Skip to main content

Full text of "شرح ہدایہ - جلد 5"

See other formats







رگ 
مہ ۸ض تگ اکتب 57ک بل 







چا نت 
- 





زیر ین ام 
4 حم ری ہیاک 


ذو 7 اور وہ 


ای 
0 ً22 
مہا 











تپ ےَ 
27 


: میں رھ هو یا 5مہ 
ین کن ٹفل یقت 


اکڈالیکہ حایس مھا یھی _ 


لان صہیربردرر اے :0147377240006 


مسج 


مدففَرضليے ےکن ارفونافیں 


اہ ٹین 
رثات بل 2013,امئئل 1۸3م 
طائع. اشاق اے ماق پنراہہر 
ستی _ ا ےم 
مت ۱ ۔ کرو ےے 
براح 
ضروری التماس : 
ارت کرام ہم نے ای بساط کے مطابی ا سکاب کے نکی میس 
پریکیش کے ہت ہم رھ یآپ اس می ںکوئی خلشی پامیں تو ادا کو گا 
کین ا درستکردیاجاے۔ادارہآ پکا ہے شک رکز ارہوگا۔ 





















مقر ررفقوںے 































نیبم ھا برافاطحد کی رعایت 7 
نی کےتفیی ف ہو نے کاتیاز .... یبیه.]] 

کتاب السکاح نا نک رن ےکا تخب ریت . 
فا تاب نا کے جیاان ٹس ہے 4 مومو 2۳۰ یرد یجنک اباحتکامیان' ى۳ 
کابفاا کی مطابشتکایان او ...لود ۲۳| مگیکود یکھج اب اریہ ... ۳٢‏ 
گفااکانیاضم.. ٣۳۰‏ فا ںاکرنے دا ل ےکی ققیلت شش اعادمش.............. ۳۴ ” 
تحریف نیا یش نا ہب اریہ .. ۴ نار شک ر نے وان ےک دگیریش احاریٹ ۳٦۰‏ 





تر نکی رش بی فا کیا اہی تکایان 07س 
اعاد کرش لمکا کی انی تکایان 
الف کے نزد یک نا نک اہی تکامیان ۔ 
ا کی شر فی تکافی یان:...ْ 
لمت ابرا ھی یل میا ں کا طریقہ وس۸ 
زا جا ایت دا شادی کےخخلف ری ے......ٰ 
()زواج البعولة... 
زوا اپرل 


ٹیا ک تجح فراہب اددال مخرب کے انگاد ........ 
فا کے ذد یچ نوا ین پراسلام کے احسانات یی 
مالک عدشرنتییان 
تتل افقیارکرنے می فۃ شا نی دن یکابیان ۔ 
ایاب وقبول کے ا ہکا مکامیان 
نا ںیل ینہ ماش کوٹ نکر نےکابیان غو تا کا 
مرے اقرارثوا عکاعدممانقبارکابیان: 
اعیاب وقول اوران ک ےت ہر نےکٹرا اکا 





























"|| شمادت ناش پابینادمتروروںکااعتپار ۳0090ھھ0ل727 
ای یکےنرک الفاظ فا اتی یان 0٣9"0۳000‏ 

۰| یجاب وقول کےصیخو نکامیان وی 
اییاب وقول کےمیخوں سے اذعقادنکا ںکابیان ۔ ۳۰" 















لویه ((ش) : : 
تا 
تمكی کردا نے الفاط سے اما دن یش ناپ اج :رٹ 
نوہ ے انا داع من ین یک دی لکایان 















یجاب دقبو لکواہوں کےروبروہوا۔ 
شہاوت لیا می ذئ اش یت .. 



























الفا ظط اح مقر نشی اع ....... ۷ شبار تلاح می جب ماق گار سیت ٠٦‏ 
جن الفاط سے اکا یل اوت .. || مپاشراوزوکیل کے پارے می ٹیا ام 


انی کے مطالن الفا انتا د لاح 
وع دنک رالفا کاگم 
نوع نے ادا ںکنتی نم ... 
لذذا ارد ےکا ےکم انظادیان 
احوال حرف سے شبادت نا کا یالنا. 
یا کےکواوٹون فی ا ام کایان 
بش ریذگواہوں سے ےی سکیا 


مک لکی مو جودگی می وکیل کے نا کشر ا ا 
شواہوں کی یجس می ہون فی انقبار 
3 ون کےذریچ نا یکر نےیئم... 
.ا بین کےذزرینا م مٹیکامکان.. 
/ ال خواہرکیتز دک میگیافو نبرا کم 8 
|۵٠,‏ دنر رت فی ہکا کے عم جازکایان 
خیرسقل ین کےنز دک لیک فون فا کے جھازکا مان .. 2 






















نکائ مم شر ڈگوہی کیٹہوت ‏ احاد رٹکیا ۰أ ایا ب رتو لکیییکا کیک ہد ےکوننی یا 7 
شہا ون لا تھا ذو ین اخلافکایان:: ۵۰ اباب :قو لکیتن س کی ش کیا ٦‏ 
میا کش یرددلا ت تلق اکا شر َضل فی بَيانِ‌الْمْخزنات می 











: شبارحفائپا لباقان سس٠‏ 7-7 یسل کرات ٹا کے پان ہے پچ 7 
یا نکی شرائش نخی بٹکابیان؛ حریات ئا وص لک خی مطابقتکامان .. ٌَّ 









گذاہو ںکی مو جودگی می پش راہب اد یع ١‏ ذفرق غی رمقلد ین کے نز دک اریم ےنکا کی اباحت وآ زادئی 
مگواہو ںی شرا ئا یس عذم دص فکامیاان.... .٥ھ‏ آ مین یا ا ا ا ا وی 


خلا حک یگواہی بر وصفت یٹیل جرا ہب ادبجہ 


فر خی رمقلدمین سے : رک لاقداویاںگاع شی کے : 
فنوس شیا می شا بین کےسات ہونےکابیان.... ۵۵ 


حرمات ابدیہ سے کا کی حمت می خی رمقلدی نکافق تن پہ ۔ 








شہادت نام رآتی لح لکایان 7 
رق داجیاری شا کےافظا دی راہب ارہ ٠‏ ۱ 
ولا یت ئکاح شی کور تکیاحقیت .. ...۵۹ | ماںاورداد یک طرف حم تکایان...۔ 2 
سیا شبازتکاقایان .....ْ ۵| محرمات نسبیہ کی تفصیل کا بسان......اے " 





اح کےازادمی شض ردرتز پان کے سو اکا ے۵ | جلبو ینوی ین ابی خا لپچ نگ یکیحرمت ...... جع 
ذئ کی شباد تکایا .۵| ریا تکوئ کر ن ےکیاقمت یل اعاریف 















فی رضات ز ضوی٭ِ(ِلمم) 
حرمات کک انوا ےک دضاع تکایان کا ا وھ 
معراحرت' تع ٹیلف وطاف کے اذا کیا 
رضائ ےک و لک تمتپاعاںکایا 
ساس اوس نکی بی کی حم تکامیان 
ساس کی جزمت وٹ ین اسلاف سے روایات 
اٹ یدک بن سے نا کیاممانعت .. 


شیا یی یکین باج یں ق عکرن انشآ را چو کے ے..... ۱ 

.دیو ںکوشیاح می شع کرن ےکی ہمانعت یڈ چیب مات ۹۰٠‏ 

ملقکی عدتکی رت یش ہ رتو لکااخیار سس ۳ 
:خورتاوزا لک خالہ پیا مق 





























اش کےنز دی کاواطت سب قرمصت یا ہے وو 

پاپ ذاداکی یداو لکاعمتکایا ن٠‏ ٣۔‏ موخول ھا پٹ 1 .۹۵ 

متوما بک تمت برا قکایان ۴۔ دک رای یھی یا مالک عمکر: 7 
.مو جناپ سے لا حکر نے وال ےکی دکیدکا ماع :........... +۸ رکفروشرگ: ٹم اس یہس 

سو گیا مال سے مکاح حم تپ اما 7 ۱ 








رضائی ماں از دض گی کی نکمم تکابیان ٦۔عدت:‏ ۱ 
نما ءا ناف کےٹز در یک رت رضاع تکایان سس ۸۴ ےجا ںگیاں: 0.00000 





حزمت رضاعع تکا تب پرقیا نک نےکامیان : 


حرمت را عت ےےتعلقٹعن نشی برا ین کایان 










8 وت 























مات دضاع فی لکایان امرس ۸ 1 ا کول 2 

زوئی رضاععت میں شماد تکا تیم إا فقو دالشوہرگورٹ سے تاج ے۹ 

ہحرممت نیا کا سیب رضاعحت دد یہ ہو ےکا یا ۳ :لا ا خردال ی کورت نس ےکا ۹4 

دوہہڑوںکوڑکاج میں ش رن کی حم تکامیان .....۔.. ۸8 ۱۴م ہیکزت ککےاصول وفرو تام ہؤں۔ یی وا 

دو ہو ںکواج یں کرنےیعمانتکایان............. ۸۵ ۱ ۱۳٢‏ عدماداشگ ی تقوت:.... 

دوہنو ںکراج میں ا کر ن ےکی خزمت لف دخ فکااجمائع ‏ | ۵ا۔ جن نکی ددس ری شای: ۸ 
.فیا م شعم اعت تع تحلقی قامدوفقیہ سا ۸4 ]۹ قد ولوکون کے ہا لا 












میلو ء ےکی مو نکی اد کا ... ا عدمقریت ددضاعت کس بت کامیان 

ولک کر ےک ت ش اماریٹ ۸۸ رہ ہک سشرو ذف تکابیان -۹9 
. نام یس دوبان یو ںکوش کن کیغ ماع تکایا ۸ زا کےذریےمرمت مصاہرتکائدت. 
: ایک :نتم ددببنوں سے فا کشم ۱ھ ۸۹ مت مصاہرت کےسات رش لکایانا۔۔ 


دنو ںکوفاح شش ت کرنے ےعلق چن تی کل ...... ۹۰آ مصاجزر تکیتحریف گمکایان 
































ے2 
وا بت کے ذر یج ما ںک ی7 خت میں فۃ شا ٥‏ کابیان خ اگیی کے مطابتن ا تاب باندی سےعدم فیا کامیان... ۲۵ 








زی جم ت مصاہرت سٹمدت نیت کدلال.......... ۱۰۶ ] ا یکنا گورقوں سےا حکااباحت کےاساب...: 
نا ےترم ت نا یں مہب اروا لن سے ۱۰۳۴ ال یکتايی ے نیا عکیاایاصت مل ماپ اللہ اہی گا 
زی سے پیداہہونے کی قرمت مش شی راب ار بر .۱۰۶| جویعورت کے ساتھ نیا حک مات کان ا 2ا 





بت پرست پا صالکورت کے سا تنا کا مم پچ 
بت پستوں وش رین نیا یمان تکاالنا 
حلت اترام مس میا ںکرنےکالأی ان مقشوعم569' 


نا سے حرممت مھماہرت خابت ضد ہو نے یو اٹل خظواپ رکا نم ہپ 
غْل زیردم وثو لکی صورت ین حمت ساس میں نراہپ 















شہوت سے تیچھونے بی و تقر تکابیان عالت اترام کے کا یں نراجب اد بجہ 
طرصت مماہرت کے ذرائع واسا بکامیان' ....... ۱۴۴| عالت اترام کےا م ٹیک بت ککاما 





سے حم تما ہر تا فابت ہن اتیج ئیات ..... ے١۱‏ 


جب انی یجس ے ہوقاعد دق ٠...‏ 





ےےہوٹی می تچلوتے وا لن ےکی حرصت مصاہرتکامان ........ *۱ أٔ لمان یا لتتاب با ندکاے نا غکرنےکابیان بک کآزاد ٠‏ 
پا ندری رۓ تلق حرمت مصاہر تکینغی جزئیات سیت ال کر ا کےا کان ... 


مطلق بیو کی عدت کے دوراع ال کی بن سے نکاحعککاگم .... 1۱ 
ایک بو نکی عدت شی دوس کی بجانع سے اکا جک یما فعت ٹں 













اکن باظلام کے ساتھدنا نکر نےکاعدم جو 1۴ 

7 زاوودں ے نیا اورکنیروں س تل ففی اظام ...... ۱۳ سی 0 ا تس ات لال 
آزا لیصحت مرک دان کا میں ےگا گن 0۵ آزادوہ نکش کرنے نف ی فا ہبکایان سس 1۳۹ 
نیی سکبحدت ون ے لغم نٹ ود یک مدجودگی س1 زازادرت نے نکمم 

پان یں پرھذزقائمکرنے مرآأتی اخ ف واخلاف آزاوکورت سے کا کر ن ےکی ایت .. 


اختدلا لکامیان آہذہب×سسمساساسا +12 ۷أ لگا کے لد پا دی کے پیدےکامم ..۔ 2 
خی رشادیی شدو پا ند کی زا لکوڈد لکامیان .. ۸ آ زادبید یک عدت کے دودا نکنتر ےکا کاعم اون ک ےگ م 








ان گکیاعدمنأتی اہب ار 
ایی سےا می جو علماء کےا تھا یکامیا 
۰ پل کاب عورت کے سا تح فا کن ےکامیالنا 

تیور نف یغرم 
یں ے :کا نی نا ہبکایائن 


عدر تگزارنے ش اہب ار یع 0و 
زاوڈ کیل ار یدیوں سےنیا بعک نےکایان تردازراح 

کےأقی ماك لکامیان 
چارےزائ نیس وی بش رطانصاف در شاک ی یدگ..۔ ۴م 
نجررازوا نے تع اسل کرت ادرجد بت زا افکار ۱۳م 





















فیوضات رضویه (نٌ) 
اجازت وپ کے خی رفا میں ن اہب اریہ .... 





















سے کی 

























: یڈ ان سام رشامندکیکام ورگ ٦.‏ ۳۴ 
روا کی ا از ت ا شس نشی نٹ یکا یا ا ا ےسا ا 
:پنرکی شاو یکرنے کےاساب نقهانات.... .۸| یکو کی امت ضرم کا اصع عب سیسات ا 
:مر کی شادی مین برائ یکا سب : ۷۹ رج می شا راغ ہنی نف وت م.... )۳۱۳۳۴ 
نیک شاد یں کےموا تفر مکرنے می پل و :..... 11۹۹ و اوت برقول ماق لکیاجاۓ؟ 7 
اق اكکرہ کے کا یع اجیارکامیالنا ۔ 7 مو سا تریس تا ضی کے خی کشر ماما کت 

.۱ نابالففی رما فک کے نکا یش اہ بخاظ ان فوکی کےا مار فا کاندتکایان... اعت 

٠‏ ری شاری ےتل لیلق رمیاوراخلا یگم کی ور کے کےانتیار کے انام می فرق ہے عت 
کرد ےنا کا اجازتکاشرلگم ۔ ۳۶۴ أ کر کےمت فا ری تی سال....ْ غ۲ 
عور تک خو زع قرکر نے میس فقش ان یکا مو خیا ریغ سےفرتت کے طلاقی نہد نےکایالنا : .۹ 




















وی کے وا ی ددسرےکااجازت کیا ینا سار امس 6 
۰ ما خی می اظہار ضا من دی وک کے ساتفای ...۱ 
کنوارید کی1 جازت کےلف رکا ں کرش 


فارطا لے ..... 
جب ہلغ میاں دی وگ ایک فو ت+جاۓے 















راہب لقھاء و و 0 9 0۳70ھ 
ذکر رکےعدم ش رط ہونےکایان .... نول ی تآڑاوکرنے والو ںکاے 





مہرذکرزکرے می أقحی فرامبکایان ولایت کےا تال ین ںان +ب ا رجہ .. 
یمر سعلومکرنےکامان پٹ سان دای ت حا ٢ش‏ ا 





وی او ا عورت کےانقیا رم رأقحی فراخجب ارب 
می دصرۂ ری وب سے پکارت زان جن ےکا ۸م ک۷ فی سد انپغلم ولا بت ٹل اجار ...' 





اح کے پارے می سن عورت وم روش اختلا کا ان سحصبات کے علادوددسم۔ ےر 


اکا گور تکوستل وت پرقیا کر نےکا ین و ای ول یرت کاخ یلوم ... : 
ناباغ ل کے پالڑکیکا نا جب دٰکراۓے ۱۳٢۵...‏ زکوکرنےوانے] قااودعا 2 فا ون 
ولانیت ناج کے مقرارو لکا ان ولا یت حا اسبا بت یکا ین 





ری گی ذضگہحتش7تآدمخماعاع 
با پکیل حدم امجازتہ نرہ برا ما کاءیالن 
چو ہگ یکی تی اوراس سے دقو لکرن 





مل کےاور اگ پش کول یت تصرف کاتن 





سو سس 7-7۰ 
























فیرضات رضویه (طِم) _ 














شع کے نیک ش رثا کے انے ےکا عکاعم ...... |٣۷۶‏ جبکورتڈ ویش ےکم کشم شادیکرنے..... ۶۷۳ , 
عورت کے ہا پ اود ےم ےکولن نا کردا ےگو؟.... ٣۴۳‏ أٔ جب ا باغ لیپا کےکاباپ ہرم مکی یائیت یکر دے آ۶۷ 
جںعورت کےاولیا ون افتکا حکرایا............ ۲۴۴۴ رٹ کی یازیاد یکرنے مس امام صاحب وصاضین 

جب برابردر ہچ وانے ددوکیوں ئے دواشخارے _' کرقرق 





9و0 ج جک شادیظاما 
کفو تما خی جز یاتکابیان شف سا ا 
کن وناج کے رق واگدوااب ٠...‏ 
تَصَل نی الَوَكَاقَۃ بائتکاج : 
لف فیا ئ مش دکات دخ رد کے جیان یل ہے پ4......٠‏ ۲9 
کات رکا فص لکن ی مطا رق تکامیان... 

ایک ینس کے ما شراو کیل ہوزےکامم .. .۶۷۷۱۰ 
٢‏ 50ل 





فک نھ لک یفخ ی مطابقتکامیان .... 
شع می لک کے اتقبا رکا یانغ.......... 
اح س ککفوییس انا مرا ہب اریہ .۔ 

فت ین چ یں کے اقبارکامیان 
عم کفاحتدکے بادودفاح 








یکو ہیں نیا حکر نے وا فور تکایان ام صا ۶85۷ مکل دم کل ک ےنام وکالت کاب نا................ت ٭ھ . 
یرس بی ہونے والے نیا میس فے یت یک اختکاقی روایات ۲۲۸| تاعدہوکاات ان چززدں میس ائہ سے چہہاں ایل مال ٠٠.‏ 
ال کےفنزد ہک نا می لکفوکا جوم .................: 1۵۱ کے دی را سام مک متصیدپوراہن وکا ہے اف 


کفوڑیاج میس اعتبار بکامیالن 
. کزات کے افقبا رم نشی اہجما ںکابیان 
سید ہکا خیرسیر ےکا کنقی مہ ,+6 : 

موالی کےکغوئاح ہو ۓکانقی .... ۵۷| آ اک امازت کےا رام کنیٹ رک یدن کر نے کات 
دن دارگی ئ شکٹوہونا۔ .تحرف کے اقرارمی فت ش اق کا خلاف .. 
یئ دید یکاتر نکد ے کاب وقو ل کا حتاف ےئ : 










تسمرك۸خض۷ مق ٹف س نی مکل سےبفی پر 




















مال کےانقبار ےکفوہو نے کاپان س ات بس.8 کید ٹر اور انی من ا 
اپ کےکفودہو نے می نأتی جزئیات : کےا ما خدا نع ۴۴ 
کغا+تکا یدارعرفد نیوکیابہ ہے :اعد تن ما وففی کم 7 .: .2 
خشالی کےانقبارےکغوہون ےکامیان: ۰۰۶| شیفون کے ذرییکا اتیل لے ساسا 9ط 
کذات مال دخرشایکو نیلم .. وضولیوںپا1َ ای ول 1ورک ایل ىےعق گرا کامیان ۲,٢‏ 
پٹ کا قیار ےکفدہونےکایان ا کا مھ جن مات ے8 









































ول کاہدایت کےخلاف پیا عکر وانےکاباان عورتکاک مب برداضی ہو نےفقق مان 902سوو1ویھئئ 
وی کاکنی کے ساتھھ نا ںکرانےکابیائ.. یں درجھم مر ہواورکحبت سے پ للا تی دے دک جا ے؟.... ۰۲ 





عرفدعاد تک ترف:......................ز 9ج1 || صحبت ےچ لطلاق د تی ےک اصورت ش۴ کایان.......... ٣۷۴۴‏ 
۶ض اقام:.. ۹| رفول ےئل طلا قکیصورت شی کے پارے مل 










یرف حا م انی مفم ۹ أ خیزبب ۵۰" 
٢رف‏ خائ یملع : رئیا شو جراگرفوت ہوجا ےو کرد کاگم ۲۹۵ 
رف شر یکانقی مم ۹| دخول ےن للا قکیصورت میس صف مر نقماکاھاغع. ٣۹۷‏ 





جبۂمپرنہذ نی ےکی ش رط ذگائ ة م ری ہدگا 
مر کے عم ذک ری سورت ‏ نی رکا نی مان 





حرف مرف طلل قکومقرکر نے۷ وی ے.. 





ےہ ارک ان ے4 ۰ |ٔ ول سے پیل طلاتی دہ سا مان دی ےکابیان: اس ۶۴۹۸ 
باب ہنی مطابقتکایان ۱ .7-۰ تل از دخول طلا قکیصورت می ودقول پراحسانکابیان... ۲۹۹ 


فو ےیک لطلاق دن پا رشرآتی زاہب َ 
دفو سے پیل اق نے حدم دجو ا پا لمکا اق <٣.‏ 
معلقخلوت ہونے کے بعد رد ین نا ہپ ار ك۳ 





















ہرد ین پرویدکائیان متام ور تکانقی مطہ وم ات نی ا ا 
* رک ذکر سای کا کے چا نکیا ٠‏ ۳۰ میال ووٹ کا یسوی مقدار بر راضی ون کایا 

ہرک ادائی ےکتلینی نر جات کابیان ند ۱۸۳| آعارکے مان وفات فاوف ے قوط کامیان۔ 

انید ےکردوتی رٹ رفقی راہب اریع. مرک عم کے ہاو جوداتا دحا ح کا م 








۳ ےمم رکیری عصودت م لگ کایان, 
مر از مقدارکایان 


خظ کے حدم کے زیاددکرنےکابیان 
ٹل شد سرپ اضانے می کوائ کی عد قرورت ۔ 





تم یمم ۷ عورت کے رکے یکھج ےکا موا ہوتا سز ھا 
ہرک مقدارٹش نا ہب ار یر .. ۸ شاو ہگ صودت یی ام ٹلا کے دک اکال ہر 














ازوایعطبراتاورسا جزاد یپ ںکاہپر ۳۸2۰ اکم و سرت کاپان مب 
ہرگامقدارہش او لہ زاب ب ار ہر لو تج شی س1آ نے وال ےگو ارت ابیان ۔ 


تم یت کےہہرہونے م لنٹ خراہب ار بعر 
پر رک مقدا رش نت ی راہب خلا شروائ لوا رام قف .....۔ ۰ 
دس ددم ےک تقر رکرےے )کم ا 





۳" 















[ فیوضات رضویه (ہلكم) 
ذیاع می نیا ریب کے انقبارمی فق شاتی دن یکااختلاف.... ۳۷٣‏ 























خلا نک کی شرط سےمشرد۔کرنے میں نراہب ارہ سی 





وب ٹپ کی مو تکابیان اکرش رط کےاختلاف کے راومہ کیا خطل فو ۳۳۵ 
تھی ہونے ‏ مب نا عکامیان ناش اخرا لکش اش زاب اریم 7 ۱ 











ایشا کےنزد یک نا فا کے ذرائ ساب 





ررش یی بل م نظ کیا جاۓ 











عورت ہعدتکاداشگی کے لازم ہے کایا سو ۳۷۴| غی رشن اشار ارت ش منکیاں۔ 
تا بالغکی عدت مش تی اخام ۳۵| اگرخرنووف چافورکیرنفریاجاے . 
٠‏ کور تکوستا عکاداشگی جب ے... ۳٦‏ یرمال کے مرن ہون انی مان ۔ 
عدت دا کے نان طحق تی اکام || معاوضہ ے دای نیز کے ہو نے می شواح واحا فکا 
ٹناب شغارکانشی مان اخلاف ا ا ا ا ا کی 





ما شفار کے مرش نی نذا ہب ار یر 

شو کی فدمت یا قرآ نکیا مو رم رکرنے بایان :... 
١‏ تی رقرآن کےہہرہونے نذا بارجب.... 
آزاد یکو قرارد نے مم أفنی خھ رجات . - 
ِ آزاد یکا نر رکر نک یکراہت می پت نقی راہب...: ۳۲۷ 
قولیت ا لمکا قراردیے ش رأئی نراہب 
عرتکام رقف یس نت ےکرنٹ9 ہرک ہرک رن کایا 


رف رموصو فکپڑڑےکود نت رکیاجاۓے 
الما شراب اخ کو تقررکرنے. 
خی مال متقوم کے عد مہ رون ےکابیا 
مرکو ہد کرد ےکایان ., 
شراب یا خی کے مپرنہ ہو ےک دش لکابیان. 
یم کا چک طف اشار رن ےکائم ...۔ 
اشاروادرا دوفو ہو لم کااخقپارے ۔ 

































ند بر رک مد دای کلف اعام. جب مشارالی ہیل ہر ین ےکاصلطاحیت مد ہو شی 2 
ال یت کن دک مہ برک نےکامیان .۳۶۴۱۰ ین فلاموں کےمرہونے م ںفقھا ء اطا فکاا خلا .... ٭د 


رو لکرنے بحدای مقدار مرک ےکابیان سس ۳۷۷| اگرفاپ فا ہدش قائیگفدگکواے سس ا8 * 
پیش ۂلہ رک جو ش نشی ڈراہ بپکاجیان.:............. ۳۷ | شا فا سرک ود فاسدہ رتا کر ےکایا : 





شحدتکابیدے بات اخدہ رض یش نل تکایان فی زی نی غمم 









تراصورت بی ہی کے پافل ہونےکایا ۳۹۰ زوین م رتف ری کاتی اسباب ٣‏ 
اع مامالنا یکر نے کابیالنا ‏ کا فاسدکی خلو تھ ےہر 800 





وگ کے اتی تصرف یر ای خرا ہب اد بعر أ ۴۳۳,٥,‏ بھ سان یلام ہد ےکا ان ..... ٥د‏ 
أ/اركل جا دیا۔مان مز کاداگی زے مںہو؟... ٣٣۳م‏ ۵۷ 
ْ نب پرکردا مہ کے بعدف لقن ٹس رس ےکوی فوت ہوجاۓ ۳۴س ۴ ۵1 
ریخ کی اورچز کے سا تح شروطکیاجاے......... ۳۳۴ ارقا کت یئل ہد خویاں ۵٢٦‏ 





پا 















( فیرضات رضویه (جلنڈگی--. 
ڑے 


متا ازیت سے شادی یکر ار کے 





مکاح کے بد لکتابت گنی اکام 
اف یکا اما مل اضافگیت الدے... 



























2 اگکتی رآ کی اجازت کے اغیرشاد یکر نےادب رآ وا 
مب رفلا موفروش تک بے کابیان ٠..‏ موجاے؟۔ ۵۰ 





رفا مک کت م پیا ییات....: 
آ7 ک کون تےالفاظاجازتشارہوں گے؟ ×كصشصصمكشذؤصص ۳۱۹۷ 
فلام کہا کاآ کیا جات پر وو ف ہونےکایان ... |۳۹١‏ 


ان کا یا عکرنے وا ہنی مر مافتا یں ۱ 
راہب ار لے و ا ا ا ای سی 1۷۴ ۱ ۱ 


کنیٹ کے نیش دو او زاس کے نٹ می فغر تق کاعم 





جب؟ تا ام طلا قش ار جو کےساتھہ تدم ۳۹۵ مپریان کی تآ قاہونےکامیان ‏ اسستشسیستت:۹4 
اور وی ۰ ۸ء اگرکوکی ٹس اپنے بی ےک یکننکےسات نک مل . 





می یرت رک اپا ران .ارت اش ۴۸ 
ا کے برکنیرکوفر یدن ےکانفی بیان 0۳۳0."ھ)) 
اگ ٹا یکنیٹرکی شادک اپ باپ کسات ھک ردے؟....... ۳۷۸۰ 
۴ یھو جنپ ہوئی قرو ریش فۃ شاف یکا تلاف .۰م 
روک زاشورت ا وش ہرک اک من جا جوول ُ 


شا کےاخیارٹی موک یکیانیتکااظبار.. 
مکی ادا کی فلام فر دض تکر نےکابیان 


۸ 


7 













تہ ل۔ 7 دو کال ھ؟. 2 ہم 
کیاشاد می فلا ایر ری رض مندریشرطے' لام۷ نی ال ےت میس ائی مدکی ضر ا 


دن کی فلا یش ج راو لا ی تکانتضی مان بس 
نام کے ری ا فد شی یکا الف .. : 
اگرکوئی 1 اکنٹرکی ماد یک ہے کے بعدا تی لکرو ھ۔ ۳۵ 
تاس ول کے و نکا یکا .... 56 ا 
متتولہ بانر یکا ب٦‏ کون کایاں..- : 
کین رکے ساتحوکز لک ا جاز تکس سے لا جا ےگ 
7ز کیا جازتکامیانر 


موی1 می سو ی2 
کااخلاف 










ملک نا دید یک1 زاوکرپ ہو پل خاوند کا زادکیاجاۓ ۳۲۵ 
۱ پیکوداپس لین کے ا ار کےمقو طکانیان سس ۴۳۵ * 










نٹ ..... ۸۸ | بَا نگاج آمُل الشْرْك ا ۴۲۴ 
ا رلک فا ایت نو5 لہ ا بپ نشین کےا کے بین ٹیل ہے ےُ 


کشر کےا کات یک مفابتتکامیان : 
: اسلاماورردادارگيٴ:۔: و 
ک فص گوا: میں کے خر پاغدت کےدورا 


زا سے لے وانےافقیا ری نیا غ اگ م...............- لس 
مکی سآ زادہونے بن فا مج أْی مرا جب ادج ...... اا۳ 
مکا کی کا م..... 












فیوضات رضویه (ملام). 
٭.:سمًِِٗپەسشیہچج مت 




















ما ئکاف رع شہاد تکازت م ری ا ام دارالاسلام می کرت دا کی عدتت پت ماحافکا شاف .. روم 
ا لکنا بگورتقال سے کا بل اجار ےکایان ..۔ اگرمیاں دی یش ےکوگی ایک رت ہوجاۓ؟ سس ور 
یٹ ک انی ال بای کے سا تھا یکر نے کے بعد مرزرپفق ‏ لیم شس ٹا 
اسلا تو لکرنا پسسیسیسسامس بے ۴۴۴۳ ۱فاو ا وو کےارقر او آف لق نی ذابپ اراقر.... 





عدت ول اسلام رفاو کے را راج ہونے ٴي اگرمیاں یوک ایک ساتحومرم ہدنے کے بحدایک ساتھ 





ال کے ہراشا مہوت رق 
انیس .۴۳۷۰ 





رھ ادے اج زوین کے ابطا لی ینتا ءا حا فکا 
اختلاف جری شادی تھا تی" 






اولا ددین کس کے تا ہوگی؟.. 
ترک تال بتکایان 
کرت لماع ہوچائے اود یکا شوپ فی سم۶ا, 
یسک شوہ رکےا سا قول شکرنے پکف اکم ...تہ 
ا نشرک سےا کی حم تکایان 0 و 
تفم بی قاشی کک ےطااتی ہونے می نقہاءاحا فکااخلاف . ٣٣۴‏ 
جب کو حودت ذاالھرب می مسلمان ہوجاۓ؟ 


مرو و وت 0۸ 
کیٹ رازوا کے درمان پا پت مک رن می نی ۱ 
ترما بیدیوں کے درمیا نیش انصاف ص898 

اڑا کے درمیان تقر ہار فی کے مطا نعل 



















عرت کے رہب بد لیے می حد ف بی کا یا ا 
وت سکع ول اسلام فی می نت ٹا ات مقر ار دو رکید کے پا چا ےکا باحت٤ا‏ ۱ 
۴ اناو ران مدکی کے ےجو ککساں ہوں ے سث ۰۳۷٢۲‏ 
رکاش یلان ےہ خماوپران رگ بار ٹیم می فت نیش یکاترول... سم ١‏ 
یدگ کا بکیاہدگا؟ داکافرقیاقرکھنا............... ۴۴۸ ازدا قش ععع لک تاءپگیدکایان ہسسسستیی ۰۴۹۵( 
اف رمیا وک یش سےکوگی ایک اسلامقو لکر لوان دونوں خانکانظاز داع رآ یق کاافتیار لم 
١‏ 


آ زاؤگورت اورک رک تقو قی می اخلاف .. 
ردپ نرئ کی ارگ ای :غام ت93 
نام رد ٍ 1 


ازوا یف پر نے جانے میتی رکامیان 


انار با رجا یال؟................: ۴۴۹ 





شڈ شر ای ےس ےپ 







































ہے ٍِ 
کی یوکیکااپنے ےکواپن سی ون کے لے یکر رضائی با کی بن ےاباحت نا کایا 






















اتی پادکی میکرنے پی۱لف دخ فکااعاغع .. ۹| رضاعتکادودھ جب پا شال جاے .... ۴۹۵ 
سیارشادکی ہےعھل ابق فٹی اھ ۴۳ |ٔ اغقلا طط رضاعت نی سا کابیان سن ۴۹۹9۵ 
تن زوحیت می گرنے کشر ہدہاش خاہبارہے .. ۴ || افرارزو جبطو راس مان سی بتف لی ہے س9 ئ۹ 

۴ اصولئع ین قرمت رضاعت 7 متن بک ظرے ...۲۹۸ 
وا تاب رضاحت کے بیالن یش ہے پچ دودھ کےکھان یں لے سے عدرم رض ععت سس ۴98 
تاب رضاخ تک انی مطابقتکایان ۳۴۰۴ اکا ام سےرضاعت م نشی اتلاف ست ۳۹۹ 
راع تگنتیمفوم دو کے دوا ئل جات ےکم : 05 ور 


تن کے مطای رضاح تکابیان ڈو کےددول جنگ ررضامت ۷00۲ی 
اعاد یٹ کے مطائ رضا عم کا یا تخلیب رضاعت م ںفقہا ءا حا فکااخاؤی ۵۰۱ 


رضاع تکیکھذ کی اورزیاد مق را رک جم یما ے سی ۴:۷4 
دررورضاعت ےا فشی غاب ابچ ... 
: تدادرناعت م نیت ید شال یکا لاف 


کنوارکیلڑکی کے دودو ے رضاع تک اگم۔ : 
عورت کے مرنے کے بعزا کا دود ڑکا نا۶ 1 ۲سپیبت 
دفات مر ضع کے پودوانے دودھ ےترضت رضاخت 

































پا مرصددددھ پلا ن ےکی رضاعت مل سی تم سب ۳٢١۸‏ 
رضاح تکیاش رگ مد تکامیان' جب رضاع تکادددہ مق کے زر یتاج جا ... 
دترضاعت مل ائی نرا ہب ار بعر 0۰" ہرد کے ود ات نے ےعرمرضا عحتکایان 
رضاعح تک اشرتی مرت کے برقم ت اتا ہل سس ۳۸۰ کرک کے دودھ ہے عدم رضاختکامیان 6۰٥‏ 
مل دود ہوا لے وت رضاعت مل انی ذاہب ی898 جب؛ڑگایدگانے ہو ثادددھ پلادیا ۵۰٥٠‏ 
۱ 7 ا .... ۴۸۳| با ای رضاعحت از داع لن دوفول بد لو ںکیمت ......... ے۵۰ 
قرمنت دضاعت متن بک طرں‌ے ...........0. ۴۸۸ أ رضاعت کے پارےم خواش نکگوائی کابیان سس 096 
تتدضاعت کرت شب پرقا کرنے شاماریٹ . ۱۸۹ شادت رضاع تکامعیاردنگرشہادت شر طزبآے ..... ۵۰۸ 
قرمت دضاعت کےےحرمتض بعر ہونے مل *أْ نقاذرضاعت کےگم م کورتکاا نار ساس 9ئ2 
مم سس سی ۴۹| شھایت رضاعحت نشی نام پکایانا......ُ 
لین النطےرمتڈ مل ے...۔ بد تک شارت رضاعت میں لق گی 
ترمت کے فینن الفصل لےےتق ہونے میس نت شلق تا 
کا خرن ین 





: رض ھا یک بن ہی با یکی بی نکی طرح سے . 








فیوضات رضویه (لمم) ھت 


مقدمہ رضویه 

الْْحمۂ لم الڈی جعل العلماء ورثةالأبیاء وخلاصة الاوباء الذین یدعو لھم 

: ملائکُ السماءٗ ء والْمُمَلكٌ فی الماءء والطیرٌ فی الھواء ٴ ۔والصلااً والسلامٌ الأْتمان 
.. الأُعمّان علی بد خُلاصة الموجودات, وشمدة مُلالة المشھودات, فی الأصفیام 
الأزکیاءء وعلی آل الطیييیٌ الأطهاِ الأنقیاءء وأصحابہ الأہرار نجوم الأقعدام 
والاهتداء .اسا بعد فیقنول العبذ إاضعیف الیٰ حرم ربه الباری :محمد لیاقت علی 
اللحدفی الرضوی البریلوی غفرلہ والوالدیه ء الساکن قریة سنتیکا من مضافات 

. بھاولنگر ۔اعلم ان الفقه اساس من سائر العلوم الدیّیة ؤاور الدنیاویۃ ۔احور شرح 
الداه باسم ”'فیرضات الرضویہ فی تشریتحایت الھدایہ“ اق دای ر ارس ا 
. النبی الکریم بت ۔ : 


نشی می نابلاط ےکی رعایتَ 

فۃیٹ یکی اکٹ مناہو ںکی ع لی عبارات ‏ نکاائمراحناف ن ےر ان وسنت سے ا تملا لیا ہے۔اان کے الفاظط یق رن 
سج یا رعایت ہے۔ سای می صاحب با امام سفن ےکانوں ےرات ت پراحادیٹ 
۱ پل کےا کی الاک رعا کا رہ ےا تپ یو سر تی شلہقا رن ۔ 
ک کرک ہیں۔ 
. اطم سے مب عسسلمفا2 ہے ای 
: کے ہوتے ہوتے تاس جائزأئیں اد یٹ رسو لپ را نکی حا فو ن ےک دمل گان ےکرھوں نے احادییث مرسلد پہ 
اف رر ٹہ 

(اعلام لین مان تم جوزی) 

0 ھت دام لم ام نمیا ہ ےا مہ سے یضویشرھترار ہے عالائکمہ ا بازے میں 
جوحدیت سے دو خر داع زیت یل ہ ےکہقہہ سے وضمواورنماز دولوں فاسد ہدتے ہیں ؛ جج بک۔قیا کا تقاضہ رید ےک 
وضو ڈو کش تن قضِ وضوہو:' یشاحف نے ا وا شر داضت ڑا 














فیوضات رضویه (طلاٹم) ہک 
راہ پک اشادے۔ ۱ 8 


"مَْ گا بنكُم ََقة کید اْرُسُو ءََالشَاذ ۔ 

زسٹین دارقطنی, کصابامطھارۃءباب فی مَارٍی فيمَنْنَمَ میڈ وَقَالِمَاوَتُسْطَُجمًا 

وَمَاَلرميَِالطيارَوفِی َلِكَ ۔موقع وزارة الأوقاف المصریْة) 

سآ ہ گا ے ا لک چا ےکہوضواو نم ز دوفو لکااعاد: ریت 

چناغعلام شا ئن ےآقییکونواقنش وضو شارکیابج :پٹ کرت یں":وقھقھة بالغ' ۔ رالدرالمختارمع 
ردالمحتاں) اور الف کاقبت گانا۔ 

اجب دہز یلیکا ےا یضر کک کرش 9 ینہآ بالگ کا ار شادے 

مَنْ اتل أوْشَرِبَ تَاببًالََامْقطرفِنمَ مُوَرِزق رَرکه اللّ (سن الترمذی, تاب 

موم رشوِ الله صلی الله علیہ زلم باب کاتجاء 'ھی الشَاِم َال اَؤیَشْرَبُ 

تَاييّاء ء موقع الإسلام) 

جن پھو لکرکھا لے زوردز اف کےا ےگ رید وذ ق نج کواڈ نےلایا سے 

عدی-ے پاک یں روز وکی حالت می بخو لکرکھانے پیےکومعاف تر ارد گیا ہے اود کا گیا ےک انل سے روز کی ٹوقاء 
ج بک تا کا تقاضاب ہ ےکردوز ٹوٹ جاۓ کیک مض دصوم پچزشنیِکھانابنا پایاگیا؛ اکر چر ال ںکاصدوربحو لکرہوا ےہ قال 
جی کے ابق امام کارب یہ کرای سے روڈ وٹ جا ےگانگرانم ]بیغ ارم نے ا پل کور وش رداءرکی بج 
سےقیا لکوٹچوڑدیا۔ 

( روز وزارکا ایکوش سے ت ےکرنارائے اورقیا کی ردے مفہ دص میس ہے اس کہ یہال اخرا لت ےکر٢)‏ 
ایاجاداےاورا ررداٹل ہو نانئیس پایا جار ہے جب کرروزوداٹل ہونے والی چیزوں(ش اکھاناپناوفیرہ) سےا غاے خارن 
جونے والی چڑزوں خلا شاب پاغانہ) ےی :کن حدیٹ می صراعت ےک اپ یکوشش ول سے ت ےکنا روزہ 
کلڑد چاے ؛چناغیضرت الو ہر مور اشعآ پک کاارش اق لکرتے ہی ںکآ پش نےفرمیاں 
'وَمَنْ اسْتقَاءَعَمْا قلَيقُضِ" ۔(سین الترمذی تاب الصُوْم عَنْ رَسُولِ الله صَلّی الله 
عَلَيْهِ َوَمَلم باب مَاجَاءٴَفِيمَنْ اسْتَقَاءَعَمْدَاءءشاملہء موقع الإسلام) 
کبس بورارادتۓ توم و مکی فا ےب 
ال حد بی ٹک مناء امام ائوفیلنے را ۓےکوکچھوڑ دیااورضی اعد پٹ لگیا۔ 











4۸۶ 
( )جا فکاکرنا ےک گرا ز کے دورا سی مک یکوعدٹ لات ہوجاتے ذس کے لے جائے ہےکہدوصف ےئل 
کرک ق سی کہ ب ججاں پل سرع وضوکرے اور دای ںآ مکرسابقہافعال پر اکرے؛ج بک تا کاتقاض یر ےکن جائزز ہو 
7 ہم ھا 7 ہگ 75 یی اپ 0 7 8 12 
اس لیک وضو کے لیے جان او رآ ا مل کیم ہے اوردوران فرا یل کی ےنماز فا سد ہو جال ہے :لگن ااف بے حد یشک بر 


ےل ا لکٹچوزد انت سی دند ارات "ايل کارفادے۔ ‏ 

"من اصَابۂ فی" َززقات فلس اَرمذی فلينَصَرِ فَلَوَضَا لین علی صا 

وَھُوَفِی دَلِكَ لَابَتَكَلم "' ۔(سنن ابنِ ماجەء تاب إِقَامَ الصّلاۃ وَالْنّة فٰيهًاء باب مَاجَاء“ 

فی الْنَاءِ عَلَی الضَلاق:شاملمہ موقع الإسلام 

ج نف سکورے سیر یا ی الھک دوراب نمازگگل جاۓ وو دلو کر ازس فو ضوکر ہے؛ کرای نماز یہن اکر ے؛ درآاں 
عالیکہال ے اک ددران ات چچی تکا ضرورتہواہو_ : ۱ 

۱ تا کا تا تہ ےک روم بلاتف بی ہرحال میں :اس وضوہو؛ جیں' اکٹ ہش جو جانا ہرعال میں ہت رقروے؛ 
یی وض وک عدت دوفوں نشرک ہے یکن چوک ند ک ےعلق حدیث رفص ل1 کی خر یق دو کنا 
ودک حالت مم کوٹ سوجا ےتوس پر وضو ز یں بجضرت اون عیا سی ری الڈننمارسول انگ سےروای تک رتے ہیں۔ 

"ام بَ مد وم رَيَمغ تمرم صلی راَِرَحَأ اك لا حَلّٹ رکم مَرَمَا 

وَلَ مت لَقَلإِتْمَالوصو لی مَ یْكَمْتسْکُکا .رستر بوداود یب 

لَارفبَاب فی الوصوعرمِنْالزع+شاملہہ موقع الإسلام) 

رسول دع رواب جدومیس خین کا خلبہ+وتااورآپ لیے لی اس لیت ؛ ھرآ پکٹڑرے ہو تے اورنمافاداکر تے اور 
ضضونفراتےء می ن ےآ بککگگ سےکش کیا ہپ نے ناذا دای وش کا :ور خال٠‏ ہآ پ سو گے تھے ؛آپ نے ارشار 
خر رووا پر ہے جولی کرو جاے۔ ۱ ۱ ۱ :. 1 

ال لیے پرنینرکو افش وضڑیں قر ادداگیااورعد یٹ پک لکرتے ہے قیا سکوچوڑ وی گیا چنا ضاحب ہرایفرماتے ہیں 

َالإِغْمَءحَدَث فی الَخْوٍَِ کُل, وَهُوَالقيَاس فی الوم إِلَاأنَاعَرَفَۂ لت 

وَالإِغمَاءٴقَوْقَه لا ۱ . : 

ببہ یٹ ہرعال میں بقل ضد ہے اور یدک بای تدچھی قا بھی ہےکہ(دہ برحال میں :اقض وضدہد) گرینرزیں 
تتھیل) کو نے حدیٹ لوم کیا اودافما ید سے بی ہے ا لے نوا پا رف کیا گا 

۱سیطر گرکوجیس استگر جاے وا ددئے قیا اس دوصو دنق یں ایوس اکا کال رے 

ےہ 








َْاسَ عَلَيْد'رمدایم 














کے پا وچ 77 ہے ہے ےہ یکر 7 
ت لن چوک کوئیں کے پارے میک خارسحاِ ائے جاتے ہیں :حظرت مطاء 
پیالناکمر نے ہیں۔ : 





عَسْبگم" ۔(طحاویشرح معانی الآثارشاملم 

ای کیھٹ بر زم مم سک کر رکیاحیداظجن زہیڑ گنیس کا پاٹ ال دہ ےکاحکم دبا؟چنا نشی کاپانی یالاگیائنکن پا 
برارآ جار ا رحب ان زی نے اکر اسودی اب سے ایک یش یدبا چا آپ نفر کا بقتا پا لال دیاےوہ 
کان ہے۔اورححضرت میس رہدکی روایت ہے ۱ 

"ا عَلًّا رضی الله عنه قالَ هی بِنْرِوَكعَتْ فِيقَا فَأَرَةَتَمَاتَثُ 

(طحاویشرح معانی الآثار:شاملع) ۰ 

حعفرتہعلی رشی اللہ عنہ نے ایک ایی ےکنومیں کے بارس میس بس میں چو گر یا قا فبا ص۷ پل ٠ل‏ 
ایگایک وکیں کے سال انآ ری ہیں اس لے ا کوچ ڈد گیا نا صاجب بدا فرات ہیں۔ ٤‏ 

"وت مَسَاْلُ ابر مَيْيّةً لی اتا الاتارِ هُوق الْقمَاسِ" ہے زھدایق) 
حا ا مار پڑنی ہیں ہک تال ھہ۔ 
(ۓ )ملعا ذات یش قا کا اضق کہ وک نمازیی فاسدنہہوہ یی ےکور تک نماز فا سر ہو یگزات 


شقن رونوں سے ہوا ہے ء ای نیس :لیکن جوککہ ع یت سے یووم ہوتا یہ مرد دک نماز ذاسدہو ای سے بحفر تع بد اڈ ری 
اما کرت وک پوارشارہے۔ 
۷ے نی نی ینکُم وو اوخ وَالکی" ۔(سشسن الرمذی: تاب الَّلا,بَ اب مَاججاء“ 
پیٹ مِنكُمْ ألرلاغلام وَالقّی؛شامله: موقع الإسلام) 


قرب پان وشن گے رہیں سا حدی ثگا نا پا کڈ دیاکیاے؛چناخچرصاحب ہدابیطراے 


یں۔ 
7 عَا٤ّتۂ‏ امْرا رَفتء مفْمرگان فی صَلاَواجنة فَمَدَث صَلاة إِنْ تَوّی لِم 
ِمَاتَی وَالْقعَارر أنْ لَتَنْمْة وَمْرَكرْلُ الشَاؤعی رَحمَة اللَُاعتَارَا بصَضِهَا عَيْث 











فیوضات رضویه (طت) 


لَاتَقْسْذء وَجْة اِلاسْیِحسَان مَارَوَيَاةوَآنَهُمِْ الْمَدَاهیر''(ھدایم 

گی وت مردکے برا ربئاس حال مم سکرددنوں ایک رازم مشنتڑک ہوں ق مردکی خھاز فاسد ہو جا ےگی: 
کرام نے حور تک امام تکیاغی تک ری تا لک ناخ یہ ےک یمر دک نماز فا یدن ہواو بجی جفزت امام شانتی علی ار کاقول 
بھی ہے شور تکیماز یرتا لک تے ہوم ےکور تکینمازفازنیس ہوک وجہا ان دو صد یت سے جج روا یتکر چچے ہی 
جکراحاد یٹٹشہوردیش سے ہے۔ 

(۸)ام درک وجے ٹیک از ڑھاے او تی ال کے جج ےکیٹڑے موک رر زی سے دا نکی نماز ہو جا ۓگ ؛قال 
کا تقاض تہ ےکنختر کی نما ہو ول صورت می نتر کی حا ت اما مکی حالت ےی ےہ نین چون رحد یٹ مش 
آ نہ ےکتضورعلی اصلو 7 والسلام نے میں الموت یں بیےکرنماز ھا کی او اکر میشی نشم نےآ پ کے تچجچکیزے 
پوکنماز تھی اس ل ےق سک چو (//دوٹ پٹ لکیاگیا:فدیۓ مل ے:٠‏ ۱ ا 
اَل ال صلی الله لم فی وی اَی ری فی بلس وَموَعَِش' ٠‏ 
(صحیح بخاریء تاب کان باب نما جُمل الِمَمْ تم بءموقع الإسلام) 
رہول اڈ نے اپ مر الموت جس بیزکرغمازیڑھائی۔ چنا صاحب برا یھ“ الڈعلیگررکرتے ہیں . 
رَيْصلَی اقم عَلّت الْقاعِدِ وَقَالَ مُحَمَد رَحمَۂ الله یَجُوزُء رَهُرَا اس لِقُزَةِ عَالِ 
لفر ومن اشن زفرکز رم اعت لتَاۂ تام لی آخر ضا 
فَاعِدا وَاَْوْمٌ عَلْقَ َيامرمدایم 


: 


اورکھڑے ہوک رما پڑ ھی دالا یلک پڑ ھن دالے کے چچچ از ہو کت ہے؛ اما مھ علیہ ال رجف مات تی ںکہ یہ انٹیل 
ا تا اہی بی ہے یکم ول سے کا اکا ےتا کی کے ڈراہ 
عدبی یہ ےک ۔جی علی اصلؤ 3 والسلام نے1 خرینماز بیٹےکر ھی :ج بک ھا ہراشا پ کے یج ےکن جے۔ 

)ماف واجب کے لے روزہشرط ے؛ ا نے روزے کے ای راف واج کیا3 : آلاقائ ٌ ہگ 
تا کا قاف تج ےکہاخطکاف واج یں روز ہکی شرطن ال جاۓ اکامام شاف کاقول ے دکیگہروڈز وفع ل مہات 
ہے !اگ راسے دو ری عبادت کے لے ش رط قراردب لا مآ اہی تل یعاد سح صجاگرو مغ 
کےا یر کان ہس ہوتا رت ماش شی ڈناب نکر ہی ںکجضو کا رشارے ۱ 

"غراف إِلَبيصِیام' .زسنن دارِقطنیءالصیام+شاملہء موقع 7ھ 
روز و کے لق راعنکا فیس ہوتا ا یک یکیچوڈرعدیے پک اگیاصاحب ایر کے ہی_ 


"چھے- ۱ ْ 


3ه 















فیوضات رضویه (یلث) ط٢4‏ ا تشریحات عدايه 





وَالضَُوْم مِنْ شَزْيِه عِنْة نَا لاف لِلشَافيیٰ رم اللَّاء وَالكَه شَرْط فی سَازر الْتَاداتِ۔ : 
مُوَبَقُول :ان الصَوْم عِبَافَةٌ وَهُوَأَمْلٌ َبَقيه لاکن مَرطَ رہ نوَلَتَ قَزلَه عَليهِ 
الصََّااةُ الام (لااغیكاف إلَاباشّری وَالْقیَاسُ فی مُفَابََة الع المقُولِ عَيْرُ کو 
تقو ۔رھدایم ٰ 
روز وا سد مر تہ 07 "مھ 
اوسر عیاد تکیش رط کی ین سن ہناگی ضورع اصف اس لا کا پفربان ےک دز کے 
کے متقاع ہی شس تا یش نکیاجاه- 
ہیں ان جی ےجنگ وں کل میس رشن یں تا کیچ وک رحد یٹ پل لک ای ہے ؛لبدانے 
بات دا و جانی ےک اطاف ک تق یہ بات بے پر اڑ کی ہے احاف عد ی ٹکوچوک تاس درا اورامام ااوعیل”' 
کےاقوال پگ لک تے ہیں ؛ حا اک شس قد رحد ی پراضنافژم لکرتت تج سکوئی وی لکرتاء احاف کے بیہاں حد یم قوف 









تو بھی ججت سے حد یٹ مر لبھی جچت ہے۔ . 





زیت یکل تق ری ف ہو ےکااتیاز 
ركٰ)ایکیوزنظظ یلگ سے ف ولب یکا سب آنے سے پل نان لع سال : 
کی لکیطر فتوجدی جا ؛نتا ءخاز ج نی ارکانات کے رفس او رٹیل ول سے دوراورسادوطور یر سا کو اورراۓ قائر 
7 کےخوکر :وا رنج کے مسا کےا عنام جانے گر یکرت تھے لیکن فقہا فراق جن کے بیہاں دقی نی ەدوز 
ماد ی ل فو اص کا رتک ا اب تنا "فق ہتفر مکی ان کے مار بی دائل ھی اور ودای 
نی قو موں اور عااقوں کےنملکلت اسملا بھی می تم وی تک وج سے وونو ید مال ے مقابلہ 
ں فق ترک یکا ہز یادوےاودافو ںکرڑش کےظابر پرجھوراور 








نی طط ب ہنس اورش لد بتک رون او 
مجیودگھی ےک مشرق کے علاقہ مل 
نبا نما کے زیادددوچپار تےءای لی تما اتناف کے یبا 











ال کےد بی مطالع اور روغ وم تفعی درف رسا یت 


ال ہنرزفی پکھولیا :ھکل نو دحد یٹ یل مو جو ذ ےک ج بآ 


مناسبت ظہہد ن ےکی بعر ہے مح دنین رص رائشد نے امام اوطیفہ رح انل کے 
اق علیہ دیکم نے فصن دجال کےککپوداودای ز ماشہ دن اور 
مات کے اوقا کی خی حمولی وس ت با ذکرفر مایق سا پت ہہ بیو می 
1 تی لم حد ی فی :) خور ینک سای از وو م۱ لکر نیہ یس اذ او کیا" 

فر کے ار ےم تا عق رتا ہز سظ3 انف لاف وف 


اي یا ےسیا وج بکوفتش را یف ا ےو ما یھر کی جیوئی ورائل کے می ر کے پارے می امام اوضیفہ رضانڈداورقادہ 












غیوضات رضریه (ط) 
کے ورمیا نکنفنگوہوت ا دہونے دد اف کیا کہکیاکوئی ادا تنج لآ ا ے؟ ایام الوعخیفہ جم اللہ نےنی ‏ جواب دی نادونۓ 
کباجب ب یداد نل1 اک کے بارے درا تکر ےکا رورت ہے۳ الام صاحب رہل نےفر با ارجم سال 
کی1 نے سے پیا سکی تار کر تے ہیں اک سال جب ن1 جا یس2 مہ اف اس ےجبد وآ ہوی۔ 
ناڈ للا فا ماوَقع عَرَفنا الحْوْل یہ وَالْحْرٰوج ینہ .(ماربفداءزکرن اسلمان) 
انتتصیلات سے یہ بات دانع ہوجای ےکرفن یکیو ولیت ادراس کےشیو کی اصل وج ا کی بی خسومیات ںاو 








زان واطرال بقرورت انی کی رعایت او ومصا کی با یت بش کی روح اورتقصدکرعایت اورنھا ہر مود بب 
چا گر بزءاقلیت کے سا منصفادروچنھ یآ زاد یکاا تر امادرتقاضا ےن سے زیادومطابقت اور مآ چگی ہے اود لس 
ایک تر تی باف تم نکا اتد دی ےکی صلاحیت ال بات ہے نس نے با طود برخطۂ مشمر کو ج بمقابلہ دوس ۔ سو 
میدن او رت بآ شاتھاءفۃیشتی بفریف کردا . ۰ 
: تال یکی بارکاد ٹل دعا و منص ضمنٹاھان 
کے با نکرد فی اصول وقو اح رکیل کی فی عطاغر ما ۔ اوران اصولوں نی جز مات اورنت سے درا ہونے والے 
ما کو طو دب افطیا کی ہمت عطاف مائے۔ 
اوران کےسا تھی بیضمروددعاکرو ٹاک الدتھالی دورحاض رکے+ختیا نکراممواصلاف فقہاء کش قزم بج لکنڑی 
اتکی لک من ےک قوش عطافرمائے۔ 
اورالٹتقالی جمارےعااء وفقتبا رک وت ہے اٹھے ا لفتوں اہ اموک نکی یکن یکین کی فو بن ۔کیو تب افارخ 
طمرع نازک نب ہے۔ائیطرر یتخب خوائ ال کم با ءوئش ناریا نصب ہے وورعا ض یی جار ے میڈیا کے 
ذد ینام یکاہ کلک درجراہتتادی فان ہو ن ےکی جسا رج لکرتے ہے ہیں حالاککرا نک یگراہی اب مل ردام ہے ہھارل 
دعا ہ کالہ تقائی ماق ماب لٹ مکی قد پان نیب فرہاۓ ۔اورگ راک نعناض رکش رو نفر بائے۔ امین ؛بج ٥‏ النبی 
الکریم تُ>وعلٰی آلە واصحابہ احمعینء 5 
محمد لیاقت علی رضوی 


_. چك سنٹیکا تحصیل وضلع بھاولنگر 














کابلا لی سابتھکایان 
لامش نہ ودالہا بر ٣‏ تی خی الر کت 





یملف جب عبادات سے فا رن ہو رت ہیں انہور ےل ٹر 
' کیاہے۔اورمعا لات ئل سب سے پیےاۃ وس ن کاب الیکا ےآ کیا کوک و ین ودنا کی عبت سے مضرا رخ ال سے 
ٍ ضز ہں ساوج اکا سےا عراش کر ےہر مدکی وی ردق اور فا کی رف رف م 1ہ 
یر پت -. 


کی کت ہیں اور 
برافاق ا6ا تر مس سے نے ۔اوراعں شف جانے کا ش ریت تل اوریع تک طرف سے ضیں ے 
0 اش یناب دنت اورا تاج اہر ہیں ۔( خایٹ بر الب دا1 مکل 
: اسان یغم 1 
سم ام تک یم, ال رج رککھت نیں :انتا ک نو می بر یا رین ا اف اط ق ام تکرنے اورع رق 
گی بنا ےکیونک ا ت او رق دوٰوں ہی تایودا در لن پیا انا اہ اصول نہ یی لاح یی مین شیع ہق نمی 
ٌ ام تکرناہراد نا پا نے بش رض ا اولتر ین مو جوا یی کےخلاف دلال ےکی ہے 
لا زی لاح می کا ار اس مقدوماہر وک نی جرد وکورت کے درسیان ہرتا ہےاوررٹ ے 


دو کے رز انز و جنی ت کان بدا ہو جاجانے_ ےنوک گناو لا ے۔ ےکر کیرب ال ے 
انکسنا الفری فسنری 


ا روم ےہ کا تاراب مپھی کان کے کیا ۱ 


ہے یقرب | اہو ادگ ہل تی سا پان“ اوہ یل مہب ہآ ر پا ہوک ال 
۱ انا مکیاہڑگا؟ 





“'اڈء رت ) 





0ھ0ھ'080*۳تل1. نے کے لیے اتال ہوح" 
ازع کے 





ہے یراس میں لانے کاخبوم پیا جات سے سال از شور 
لگا تلم توف مد ےم مل ےی وی لن شش ہیے: 
کاکفزف یا از '(النساء:۲۵) 

٠‏ نام ان خواشین کےک رس 7 2 کر لفظ ذیاح کے 


ھی عق یش 
ا الد ےک سا لت رن ہی رے۔ 








فیوضات رضویه (لشم) رس 
می اِقًا بَلَقُوا الگا (النساء )٦:‏ 
یہاں ہ ککہدولوک ناج ( اع ر) کک جاہیں' یہاں اس بات پر سب کا اتاقی ہ ےکا نے مراررل 


ے۔ : 
علامہ بدرالد من کن فی علال رج کھت ہیں :رح اسبیجایی' یس ہہ با ۰رہ سے ۔لخت یں نکا ںکامطلب 
مطلق ئئ ( کی ےکر )ےج شریعت مم پخصی شر کے راوکیاانے دالاعظ ذکا لات اے۔ 
۱ (البنام یشرع اابداب نہ ض٣‏ قامیطان) 
تح الاسلاسفرماتے ہیں: وا 'شرتی قد کے ہیں اودائش کے ذر لیت وی مرا اد جا ہے۔زیاد ہن راے یہ :ا ے 
مراوتقیقت ژش لی ہوقی ےکی و یکر م یچ مکرن ام تقیقت کےانتبارسے پیا جا اہ او بے 
ماوع ہوگا اح سے م اد یقت میں عقزکی لیا جاسکتا ایا صورت م اط مغ کوٹ اورعقد دونوں معالی کے لے 
مرک ماناپڈ ےگا اور جات ایل کےقلاف ے۔ 
تحرف نیا شی ز راہب ارلعہ 
یں ا یا ا و ا لے ٰ 
کا ماک :ناد یاے۔اورائ کا مطلب ہہ ےکسا ےدوخائ نأ رص یفص حضو ےل اص لکر نے تق رگتاے۔ ٰ 
لح نت اف نے بیکھا ےک کوک تک اک نادیا ا ےی ےکا ےک لا صر فو 
امنیس بینم کے ام اعضا ء تل حا لک رن ےکی ہے۔ ' 
فتہا رشوافخ می فی نے نا نکیتھریف یو ںکی س کا ایک محا یہ ہے نس می وکا یا تو ینس کے ہر ھکر 
تع لکیا ات ہے اراس سے ماشر تک ککیت عامل ہواورٹرشی ا سے بےہدل ہک کییھ بر ےتا 
حائگ لکرے۔ 
فتہاء الک ی کت ہی کنا ای کین یلت نر جصہد جہ 
جات ہے۔او را ںکام می قبت واج ب الیل ہوگی۔ : 
ہا ءا کچ ہیں واج مخت استوا کین ایک محا لہ ہے بس می انا مات وت ”ا لکیاجاڑے 7 
ا ماخ ےم وفتہاءنے بیبا نکی کیم دو خوفٹ وص لکرناہے۔(خا ہب ارب ت“'ٴ٘ل۴؛اوقاف ماب ) 
قرآ نکی ر نی یں میا کا ای تکامانا 
کت رن مآ لزا بی لی نکراک مات ا نشار َقِْیٴوَقْك 

















[ فیوضات رضویه (لٹن) 


وَرع فان جن رت مَامََگث لبَمَنْكُمْ ذِكَ آذتی ال نمور 
(النساء سس 
جس موا و وت یں ددءدو اورقین ءتن 


اداد ار پل راگرڈروکردوبیجیو لکوبرابر کو مو ایک کرد ایی جن ےت بیو وت 
0+ کال ان ) 


2 وو رر رڈ 


مم اه قرِِضَة ضف مَا قَرَضْتُمْ 
موا یقت نگ و تر رب ری وَلّا تَنْسَوا ۱ 
الَضلبَيَكُم اق الله يِما تعمَلوْيَبَِيْر ۔زالقركء۲۳۵) 
اراگرت نے عودتو ںکوبےہچھوے طلاقی دے دی اوران کے لے ہوم رمق ررکر گے تھے تا ھا ا کا1 رعاواجب ے 
گر پکیگو رج بیو دیں۔ یادوذیادددے۔ جس کے پاتھ می فا عکیگر و ہے اور اےمرد مہا راز یادود ین یر گا کے 
ذریگت ےار بس میس ایک دو ےپراا کول دک انار ےکا مک ے۔ 
۱ (٣وَبْمَلُوا‏ الیعلەلی تی ِه تلَمُواالسگاع رن تسم رُْت َاذکی لَيْهم 
اَنْوَالهُم وَلَانَأكلوْهَا :ِسْرَاَ یدارا ان کرو وَمن گان عَيّ کليْستَليف وَمَنْ کات 
: فیا قَاْأَكل بالْمنرُزْفِ قَِدَا تلم لغ أنْوَلهْم فَاْھڈز لِم وَكَفٰی باللهِ 
حَيًِا ۔زالنسا۰٦)‏ : 
ویو ںکوز مات رہو یہاںت کک جب دہ لیا کے قال ہوں اکر ا نکی ویک دیو ان کے مال یل پر 
کردواورائیل نرکھا ود سے نے وکراوراسن جلدئی شی لک کی پڑے نہہوجا یں اور ھے حاجت نہددہبچتار سے اور جوحاجت منر 
ہودوپقرمناس بکھاۓ پھر جب تم ان کے مال ایس سروک وق ارگوا وکرلوادرالکائی سے ساب لیکو 
اعاد بی کی ر نی می نیا کیا ااحیتکایان 
."امام یع الرص اتی سن کے !ات ھت ہیں رت جار شی الع سے زدایت ےک ہب ی کی ال علی لم 
نےفربا ا کیثودت سےا کے دب اس کے مال اود لک شواصورتی کی شج ے ثکا کیا جاتا ہےل تم دیندار کور تکواح ک 
لیے افقیارکرو۔ پھر ما یہار دوفو ات ا کآ مود ہول سا باب می کوف بن ما لک ہا کش اشنم ر:اوراسیر 
ےاگیاردایت ہےکحد یٹ جا تا ہے۔(جائع تر یہن الد یث ۷۷ےا مف۴) ۱ 








فیوضات رضویه (جٌم) 

8 3 رت ابو ہرس ری ار کے ہیں کرسول انڈی ال علیہ ںیلم نے فی شادل کے لےعور‎ )٣( 
چائی ہیں ء مال :نب فواصورثی ءدین: تھے :یندا رو حاص لکرنا چان (لگرق نہ مانے ) ق تر دوفول باج اک آلوزہوں‎ 
: کے۔( ہج بفاری ٣۳ء مال یثٹ۸۲)‎ 

(۴)امام یفاک ذ سکم انی اناد ناو ےر یں رت الین سو دی ال ہک یکر لکرم 
می ا علیہ یلم نے فر پا یاکہاے جذائوں کےگر وو ات بی نے چٹ س میا معت کے لوا مات (لڑنی بیو جو ںک لق ار رارا 
تر) کا استکاعت کھت ہہ چا ےکر :وا نکر ن یکا حکر اریہ اتا ہاور کیہ توف رک 
ے( ئا کے ےپ ود تک طزف نظ ٹس وق ا رانا را مکاری سے پچاے ۹ اور مر جھا کے 
لان ما کی سط۶ حت ندرکتا ہو ءاسے ناس ےکردہ روز ے رک کوک روز ہ رکنا انل کے لے فص یکر ےکا فائند ود ےگا لن 
۱ ج لم شی ہد جانے ےی چا ضر ہوچاج ہے ایر روز د رن ےکھیجٹسی پچا ٹم ہو جا ہے( ہار سم ) 
...ا خطابخام کر یی یکر لی ال لے جوانو ںکوفا کی خیب دلاتے ہوے اکا کے ددبڑے لاتدے “ 
۱ اٹ یاۓ ںای یک انا ا نکرنے ہے اش وو کی طرض یک سے پا ےار درک طرف تا کام ے 

تفوظار تا ے_ 

(۴)اام تی خی ار ای مند کے ات کت یں نقرت ابوالوب زشی ا عنسےدردایت ےک دوفرماتے ہی ںک 
نل ایل اللہ رڈلم نے فریایار تز زی انیاءکی ختوں جس سے ہیں + ا وکنا ہط لگا نا موا ککرناء اود ڈیا جحکرہا۔ 
اس ہاب میں حعظر تعانق بان ء این ود جا نکش خمہداولہ بن عھر جار اور اف ےگ ردایت ہے حد یٹ اہ وب 7 






7 





٠‏ ریب ہے۔(جائع فی ول الد یٹ ۸۸۶ےا م فوع 
۱ (۵) حضرت ابو بریورنشی ابشرعنہ ت ردایت ےک دسول ال ال یہد لہ زلم نے فرمایاج ہیں ایانس ح۷ 
پا کین کاو ین واخلا تی ہیں پند وق اس ےنا حکرداگر ایا کیا زین مل ف نب پا جا ۓےگااوکہتضاوہوگا_ 
(بائع تنری رز افریتد۱۰۸۴ءمفوخں) 
)١(‏ حفرت ابوحاتم رب سے روایت ےک ہرسول انی ای علیہ وآ لہ یلم نے فرب کہ بٹھارے پا ایاھک ۓے 
بس کے د بین اوراغلڑ لوم پن کر تے وق اس سے کا کرو ۔ اگ رالیا شکرو گے زین یس فقنرادرفسادہوگاچھاب نے ہر کیایا 
رصول کی الشرعلیہ لیم گر چو لس یکیوں نف گرا کی ددارگ اوراخلا کو ین دکرتے بواسی سے ما 
کرو الا ط تج فراے حدی اض قرب سے (جاع کا کالدیٹہ ۵۰ فا) 
ای فقہ کےن: یک نیا حکی ایی تکامیان 
حضر تع بداولہ ین عباس زشی ایڈئاف مات ہی ںیم یں سے بہتر دو کیو ا ذیادہ ہوں۔٠‏ 


سے 











فیرضات رضویه (لثم) 





علامہ حصکفی حنفی علیہ الرحمہ لکھۃ میں الین لنا عبادة شرعت من عھد آدم:ٌ ۱ 
علیه السلام الی'الآنْ ٹم تسعمر فی الجنقالاالنکاح والایمان (درمختار کتابٰ ْ 


النکاج) ےکا و 
: کی عادت یئل جونتر تدم لی الام کے زہانے سے ےک رآ حضش روم ہداو جنت ج بھی باقی رے : 
عوائۓ نکا أورا مان ے۷ :. ۰ 


نا نکش رت حقیتکائنپی میان: 25 
علار لا الد ۶ صن تقاعیا کی یں اعت لکی حات می شی شود کا بہت زیادو خی وپ (نام:) 7 
از وقہ پرقدرتگی ہو ا شک ط دوہ ےکا کرنے پراڑارہنا گناو ہے اوراگرتمام ےنا اتا تہ 
تی کم او دا لہدالقصود رابک اےگاو ال ت اتا ےہ ور ا نہیں ۔ ۱ ۱ 
شجو تکاخلبہ ہ ےک رثکا نرکر ےت ماذ اڈ ان یشرزنا ہے اود فقکی قدرت رکتا ہوق لیا واجب۔ لوٹی بی شی - 
ہر تک رف ٹن سے ررکی مایا اللہ اتجدےکام لاہ ےگا گا واجب ہے۔ رشن ہوا کرنے 
می زناواٹ ہو جا ۓگا نو فی ےکا ں کرے۔اگر بیاند یر ےکہاں کر پان نفقہنددے ےگا ما جوضردری پا یں یں 
ان کو دا نکر گا ت دہ ہے اوران پان لقن ۶ھ نیا ح کنا تراممگ را بہرعال ہوجا ےگا اح اوراس ےق لارا 
کرنے میس اوراولا کی تربیت میس شفول رہن ول فو سے بہترہے۔( درا ہکتاب اکا ) 
ما اکا حضیتکیان - ۱ ۱ 
زع میک کے منا بن اک ا ای صورت مل فرش ہوتاہے ج بکیٹی پان ا ددجہذااب وک یۂکائ شک ن ےکی 
صورت بل زنا بس بل ہو چان اشن ہوادر بیوئی کے مہ رپ اورال کےےلفقہپرقدرت عاصل نہ ہواور یخوف نوک وی ے 
اھ پچھا سو کک ےکی ما ال کےس اتلم ز دی کارتا وہوگا ۱ 
2 ٹیا نکر لصورتل اجب :چان ےج بک" یچا نکافلموگرال دجگاخلبن+وگ. زا شبتلا ہو ہا ےکا 
ین ہو نز ری ارا ای یقرت رکا ہواودہیدئی پل کن غےکاخوف ت ہو اکر ری نس نی یچا ن‌کا خلرِ ہوگرووراور . 
اماک اخراجا تک ادائی پہقادرز ہوقالیصورت اگردہ فا کر ےل اس ہیں ہوگا ج بلبراورظت پقاررنش 
کا جا نکی صودت ا دکنے ےگناوگارہوناے۔ : ۱ : 
۱ اکا کی حاامت یں ا ںکریا سز مز دوہ اختا لک حالت سے مراد یہہ ےکی ہیا ن کاب ن ہشن وی 
کے ار پا قرت :امم تل ذدرترگتا بواو رہ لقرکی اداشی بھی قاورہو یز انس اصعورت شی مکاح نکر مو الا اکا رہوتا۔ 











ا یل اک ری سوا جا تکا خوف ہوک م۷ 
ا چو بہت براو رت ےا لن دل کرو ںواگ سرت ناک ناکود ے 

ئا نکر ا صورت می قرام ےہ نی شک رنےکاقین مین اکس یٹس و لے چ 
یکا سے موک کے اتھاچ لوک دو کرت جک اس پر رک طرف ‏ یٹک :اگ لچ یج ےا ایی و اتائل 
لا حکرنا ال کے لے ترام ہوگاں 

سیل ےمعلوم مو لثرلجتے نے للا ک بادے کلف عا لا کی رعاز ت ری 
کدف بو اتا یٹ میں وایبا اوس میں نت م یہو سے 
یں تام ہو جا ایام کو ا ےکہ وہای صورت ےہا این کت جوا کی ات کے خطال ہو 

ما قرٹھی رص ہافہتھالی کے ہیں ون جوشاد یکر ےکی طاقت رک و اور 
اوردین مل ضر ونتضما یکا اتر یڈ ادا قمان ت شا ال 


۱ 
۱ 
اختلافکیش ۓ_ ٦ے‏ : نر 
۱ 











اورمرداووً کی رحح را تھا نی نے اتی اب الا نصافف "ہی کیا جگہ نے را کام جیپ ن ےکاخ نشہ ہوا ےی 


ےس سش 

ا حکر اواب ہے ال میس ایک می قول ےکوی دراو اوریہاں پرحنت مت مرادزناۓے اور بھی بجی ,اور رک 
کہ وت ات می پے نے کوال ھن ت کت ہیں۔ ٌ 

دم :ای ہت مراد ہ ےک اے اپ ےآ پ ول کا مل پ نے کا خدشہ وجب اسے نیلم ہو یا کاتگوان ہوک و جال 
ٹل پا جا ۓگا۔(الانصاف :کاب اللائ ادکام الیکاح) : 
لت ابر یھی میں ماک مل ریقہ 
١‏ ولا دا ال اوریلت ادا ھی یں کا نکی یسور تٹ کہم ردوگور ۳ یں کے بڑ ےی ہوکراپنے اپ 
ادالٰ نا پر لے تاداس کے بعرد رت ودرا ایک اھ گار ے کال پاباج قادریر 
فا لیک یا وس مان مرد کے ذ مداج بکردیا جات تمہ جوداداگردیاکرتا تھا 

رسولی پیل اض علیہ طیلم نے نیا کی اس لم یم او رق ہکا رکا کیو ںکدوطرِقہفطرکی ور پرموالات 
کے :دن ےکامناسب طف ریقہقھاءالہتآپ نے زاندالی فضائل میا نکرن ےکی بجائۓے خداتق یک ریف دا کے ٘ رر 
در ےکا شر کیا سو یس ہے٠‏ ائی ت ری نکائ یل تضورعلیہ للا مکی طرف سے ایور 


ہیآ پ کے پا اوطالب تےاورتفرت مد بی کے وکیل ان کے پچا رون اسدتےاوٹی انف یٹور رہوۓ ہے 
بہئنسےے 








اہلام 




















حر تر 3 2 : سرد ن 
اواو داس انل پ جب دسالہجاعطلیتکا عبدمساطا :وا اس دورری حا شرہ کے اندریشرابیاں پیداہوگنیں او رتو لی < 
الرخاےے: لم نے ان یں فی الا گر وی پ نے یرف نا کی ایت کی اور دوس کی رف کا کو سان سے 
آ سان 2ک دبا تا نم یب ست یبآ د بھی بے نان ددرے اع کے زیر ×۰ .بر ےکووکردارکی طاظت عاصل ہوتی 
وو ر7 








اپ ےآ زاوقی شس میں گور کی عزت 


ے۔ 


ا 





ل میس بی اکمبمردانک یا مت جو رن کا الیک :تا بحوات ( نوا وند ونام سے مرادم ردکا 
تھا۔ اش می لور کی میشیت عاسم مال ومتا ‏ جیسی ہہ 





ہو ںکا] مو سے 7211 " دوسرے سے بدل لیت اور 


خر تت بک ضرورتے ہوئی یر اش دوسرتٹ وی بن دآ نے 
ھی یسب یو پاجا۔ 





گی اس سے او 











مربپ ات شی ے۴ ہو جاحای 





سوب ہوکی۔ یظر بے 


اح الضغر : ۰ 

















فیوضات رضویه ( ەٴ مب 
کیکککیت ہو جا ٹس اوردہ چا تا نوا ہے ےت انمت تس یں 
دےدیا۔ یں ایک آ زاود تنا کرک جال ا امک درا یجاب قو لیاضردرت ں : 
ا شغار 
ا ہا تقر ے والیلر کا یا یٹس سے ا شرط کردا کرد 
سی ٹین وی ردکا ئا اس ےکرال ےگا انیج بھی مت کر ض رودبی نا سلا نے اک کیب مامت فرادلں - 
. لیا الاستیفاب ۱ 
اک نرواٹھائے کے لیےکوزت مرن ےکا ہائ۔ مرادی ےک ا۲ن اپ ہد کک دوسرے توبصورت مرد کے راتھ 
ازدوااقی زندگیگز ارنے کے ین دا اورخوداس ئا لگ رجہ را سکیل خواصورت پا ہواورجب الا ول ارہ جاتا 
تود ور ت پھر اپے شے ہرکے پا لآ جال ی۔ 





انی ما رئ۔ ا کا مطلب ہیر ےکانق یبا لآ دی ایک می خورت کے لے ہوتے اود راک اس سے مباشرتکرتاود 
جب اس کے نول ذگی ون سپ کول ار دداشوری لی دش کےا جا رد تے چااق(اپنرکر لا جا3) 


اےکہت یکس ہے یت اہ اودا پش کواں ے الا کر کی اجازت ض وت یگھا۔ ٠‏ 
ا البغایا 
یا حغعورتوں ینتک ؛ یی مکاح رہط سے تا جتا ےگ راس میس دوفرقی تھے ایک یکا ین وش سے زیادہافراوگی 
ہو کت جھےجی کاخ رہیذ مم دیں سے زیادہ نہ ہدتے تھے دوس رے پےکان مردوں سے پینسوبکرناعور ت کال برا 


کام ہھاھا- 
مور وط ریت ےواج ہے راودا ہو ےید تک شا ایت ممیت مل حطر اخ ے 


خریرااوز بی با٣‏ ھا۔() : مار شر کے انفاری ماب الکائء .15۰ .182 : ۶(9)نارگ :کاب الگا :5 

170. آم 094ب :(۳)اوداتوں ان تاب اطات+281 2ت 2272 ب(م اتل , لضن کبری. :7 

2110ی من کھبری.0٦1‏ تی ال1 26آ ن:120 : (ع) نشی الا ام اترآن. 
۱ 120 : 9)(اسلام میں خاشن 7ت٤‏ ۱ 


:7 نکی ایت می الات ف لد : ا می ا 
ا نیش یصرف وواترادکا ہیں نین شی ض رت یکیو انا ضرف اک دا ال ہیں 
7 ھے 














[ فیوضات رضویه (طلخ) 


ہے پہ بی متاشرانسائی کے وجود رقا کا ایک ڈیا مو نبھی سے اورشری نق نظ رسے ایک نا وو 0 
لابا کی یت درا کیا اد ضرورت ارز ول ے لی اتا ےکر ؟ د2ا یرالسلام کےوقت سےشراجعت 
ری( صلی 1ض علیہولم) ہ ککوئ؛ شی تن لگز ری ہے جونکاح سے خای رىی ہواسی لے علا کھصت ج کہا یکوئی عبات 
نہیں ہے جو ضر تک دم علیالسلام سے نل ےکرا بک کش وع ہواور < نت ی بھی باتی ر ہے سوا کا اوران کے چنامچ ہر 
شرلیت یل مرددگور تک اتا ایک نا ال معاہدہ کت شرو رر اہ اوراقیرال معاہرہ کے مردوکور تکایا بھی اتا سی بھی 
شرییت مہب نے جا تقایل دیا ہے پا ال بیشمردد ‏ کرام کی “ابد ہک ی تو رت لف رج ہیں اورال کے شر وا ظکام شش 
تفیرجدل ہوتادباے- چنا ناس بارے مس اسلام نے جوشرا: اعت رگ یں جوا امب یراع ضوا اٹ سے 
ہیں اس اب سےا نکی ابقداء ہورتی ے_ ۱ 
یا کےٹو ان فاتکابیان 

نا اب ے ناو مرش چو ام لہ تام دی را دی ایس پچ تصرش 
فارےاودیھی ہیں جنکو پا نبروں می ا ط رم یا نکیا جاسکتاے۔ : 

1 ا ئک لے سے با نک ہجام ے نی ان اما نک اخ گی کایک ا یز مم پر 
سو نکی اط نہب واطلاقی کیل شرافت وانساضی تک یچھی سار پنیا ڈالے :ےگ نی نکر اکر جب ا ںکوجائز 
رای ے کون جاجا تو ریہ پا بنداعتقدال ہوچاتا ہاو ظا ہر ےک جائزذر یضرف ای ہکا ے_ 

2۔ ا رن سے ایاگ ٹھرستا جج نان دا یکا رام متا کھ ریو زخدگی میں کون والمینا نکی خیب مل ے 
اوھ ریو گی کےا الین وسکون کے ذ ریرحت اضسا یکیکل کے ہر وڈ اراتا ا : 

۹ اک رید ےکہبھتا ےج کا وجرے انان اپآ پ وط رتو ںکرتا ےاورماشر دی 
پا تقولی ومفادات کےجغنا کے لن اپنا قب داب قافو رتا ے۔ ۱ 

4 حکرنے یس اہر کا عادنی ہوتا ےیگ ہار اور ای وعيا ل خ گی وگاہداشت اورا نکی وش و 
پہداشت کےسلسلرمش جدوجھدکرن پل ے ا سمل جدجدکا نی ہوتا ےک سان بی اور پر دا یک کی ری نے و 
تاس جوا کے لے دا یلد پئ نٹ ارد کے دو تی نکی “و وت اعت جو ما یئز 


بتاے۔ 

















5۔ زا سےذریسا وب تد‌اولاد پوابولی ۱ ابر ےک نی کا زنک سب سےرں یس ایال 
صا ونیک اولادیی ہوقی ےش کی بج چرے و ضرق نس کون واحیَان اورزت ںیک ناک یکی دوات حاص لکرع 


ہے پا اافروئی طوز یکو یلاع ساد اص رارمات۔ نے وخ 












فیوضات رضویه (جمم) سے ۳ 
٠‏ رت ماب کے اندے یلکن پچ چنال یبھی ہیں جوڑیا کی وہ ےپھ لوکوں کے فان ذکی کااش ئن 
انی ںاو نہیں ا کی7 فا ٹکیا جا سے چن کیج ٹر وں ما ریا نکیا جاسکاج- : 

1 طلبعلال ے ماج ہونا نز ا نک نکی یی ے چچککیگ ہار ضرددیات لات ہو چائی یں :اور را گر 
بن بر جج ہیں اس لے عا لور پطلب لال یں دوذوق بای رتا جاک بجر دوتھازندی شر ہتاے۔ 

2ے تزاماسو ریز یادقی ہویش جب وی کے جانے او ہال بچوں کے ہوجانے کی بر ےضرددیات نگ بح بل 
یتو یسا اوقات اتی زن دک یکا جودمعار برق راد کے کے لے تراما مور کےا راب کک ےگر یکا سکیا جات ےئ کا تج یکنا 
ےک ہت ہتہذ جن پل سے علای وترا یی اھ اتی ہاور او کرام چز: وںکواخقیاگرلیاجاءاے- 

3 عورتوں ک تقو نکی ادا گی می سکوتای ہونا۔اسلام نے وق ںکوجو جلند الا قذقی عطا سے ہیں :ان میس پیگی کے ساتھ 
یو سلرک اوبنسن ضواشرت کا ایک نا دج ےکن بہ تک لوگ ہیں جو یئ کے تقو اھ کر تے ہوں ڑسے 
جوئکہ بیو یکو زم رس ت لیا جاتا ہے انل لے عورقوں ک ےو قکی پا مکی اوران کےساتحد بر ےسلوک دمت پوپجٹی ایک زا ی معالہ 
سے ز یا رکٹ حیقی یں رکتا الاک چیک اضالٰاورسیا شر بدا اق ہیں سے پیٹرا لور یب ےگ ناک حال 
ہاورال سے دن ودنیادوو ںکانتصان ہوتاۓے۔ ۱ 1 

.ور ںکی جد گی پر شرکرن حا طور پیٹو ہر چون ہاپنےآ پک وکس ب77 رھت سے اس لئ گر وٹ کی طرف سے 

راس یھی پداتی ہو کون قابل برداشن جال ہےا ور کاد“ ان پت سےفورا وٹ جاناے۔“ 
۰ چو غزر تکی ذات سے لیف اٹھانا ورس ای ہوتی ہیں جوابی بات دبداظال گی وج سے اپے شو رو کے 
ایت ینان کا ایک تعیب بن اتی یں ا کی ود ےکی حول خیروواراوز گی یلکن واطرا بیز 


بین جایے۔ . ۱ 

دی وی :کے ہز ایک یہت ہیں جاک نگ اتا اد 

: دی وں سے سن و شرت کے مات اپ زگ در فرردکھت ہو ج بک ھا لب ےتا 
بی بچوں اور ا زکے ہگاموں اورمع یں یپ ری زنگ نل و ےیل جو جائی نج نٹ کا تی ہوتاےک ہن2 

اوت اع کا یالر تا ے دق ال ادای پر شوہ پان سے +ِ 

اح کے ان فو اد وآ فا تسا ہن رکوکراب ےک گر نوں اٹل ہوں قد و فات ارہ یرایریتوں خی 

: ک۳ کے ہل ہو سم ا 

ےاوردوریطرف نا عکرنے سے نت ن۔ نے عو کی بت ھی ہوگاوا سودت شی ما 
ہت ےاوردوص ری طرف ا یڑ کک : 
رہ می باہو جا زادنا کرت "ا ب زگ پھر نے 


8 ۰ 


کی ری نت ہت دی ما ےکی اک را نی کر ےا 
پک 


8 














فیوضات رضویه (طِمم) 

ےکہیں زیادود بی ختصا نکایاث ہے_ 
یا ںحکمرنے ےکامستحبطریقہ 

1 علاضی ہونا۔ 2 کا سے پیلے خطبہ بڑھن گی سا خل ہو 3 ریس ہوا۔ پ جع کے ون۔5 گوا -- 
سرانے۔ ا حور تگھ روتصب مالی 1ع زت نر ےکم وا 7 چا لن اوراخلاقی دق کی د جال میں شی ہو(ذرفتار) 
حدیٹاٹل ے" زجوسیاعورت سے ہو رانک کزت کے یا کرےء اٹ (عزرقل) اگیزآےی خی زیاد یکر پگ اود کی 
غورت ےأ سی کے مالی کے سب نکا مک گا ءانشد تا لی نک اتی بڑھا ےگا ادراس کےسب کے سب نیا حکر یکا تق می کے 
کین پن شی یادلی فرما ۓگااور جال لے نا حر ےکہ اد رذگ نے اور پاکدائشی حاصل ہو یا صلہر مک ےتذ ار 
ع۶ ول اس مرد کے یا لکورت شس برک ت د ےگا اورگورت کے لے مرد شس - 

(روا اطم انی عن الس نشی افرتھالی حرکزان شس 

علامدائکن عاد بن شا نشی علی ال رح کھت ہیں ۱ 

2 ے نیا حکرنا ہوڈ ےکی ممتعور تکوش غکردکھوا نے اور عادت وا وا وسلیقہ وط رہکی خوب جار کر گن ےک حر 
خراباں ہبی ۔کنواریورتہ سےاورشس سے اولا دزیادہ ہون ےکی ہوا ںکرن 2 ہین دہ اور ہق اورڑاتے 
ہے کا ترک رنامپھر۔ ۱ 

عورت مکوچاپچےکمرددیندار خو نی ا درہگی سے ایا کرے عق بدکاد یں ۔ادد بیگ چا بل 
انی جوان لک یکابوڑھے سے تا حکردے- 

یپ قبا تب نوا بیان ہوئے گر ال کے خلاف اکا ہوگاج ببھیا ہو جات ۓگا۔ اباب وقیول شی مل ایک کیے میس 
نے اپنےکا ری زوجیت یش دیا۔ دوسرا یٹ نے قو لکیا۔ یا کے رن ہیں۔ چپ جو سے دہ یجاب ہے اور اس کے 

جواب یش دوسرے کے الفا ظط طول کپ ہیں ۔ کی در کور تکاطرف سے ا یجاب ہوا رہ کی طرف سےقو گل پلہ نل 
کال ٹابھی کت سے 

جسبکولشی وا کر اہ تو ومردہو باعوزت نو چا ےکا کیا دسینے سے پیل ایک ددسرے کے عالا تک اور 
عمادات واطوارکی خوب !کی طرح کی جا ےت کہالما نرہ وک بحد ج کوگ ا سزسعل ہو جوطیدت وناج سکخلاف ہدنگ 
اج ےز وان کےدرمیان :حا وکتیدیکاباحثٹ من جاے- 

سب ہ ےک گر ظز زت ؛تصب اود مال می ہو اود ےکم ہواودا خلاق وعادات شی لی نآ راپ ان جال اور 
تی یں خاونرے زی دو ہواوزمرد کے لئ یھی مسفون ہ ےکروو شس گورت سے نا کناچا ہت ہے ال لکالکاح سے پیل دک * 
ےریہ لقن ہوک .ر۶1 مک نام دوںگاے متظور ہو جا ۓگا۔(رفقار اباف۴) 


نان 














فیوضات رضویه ( ملا م6 ۱ 
صتب ےک متا کا اعلا نکیا جا ۓےگا امیا کینٹس اعلاشیطود برمنعقدکی جاۓ ننس مل دولول طرف ے ان 
واصہاب نی زپننل علاء سلاجھینش ریک ہوں ای ط رخ بیجھی تب ےک ہنا با والا تیک بنت دصان ہواورگواہوارل 
بپیڑگاروں۔ 
یتکور نکی اباحتکابیان 
اما ت نمی علیہال رای لد کے ت کھت ہیں حعرتمغیر بن شع سے ردایت ہ ےکمانبوں نے ایک گور تکوٹا ۷ 
پا دا لیس نیل الش علیہ لہ یلم نے ف مایا سے دکواو۔ ہار یع تکوقائم رن کے ےی زیادومطاسب ے۔' 
انس باب مھ بین لہ عابرہ الس ؛ وید اوہ یرہ بھی روایت سے بعد یٹ صن ہے ۔ لس غلاء نے اک عدیٹ 
کےمطا اق فا کن ور تک دی نا پا مکی الکو یھن مس کوئی حرج نی نین ا کاکوئی ایا عضو نہد سج کو ھا 
نترام ہہو۔امام امہ اوراسحات یکا میقول ہے رسول انڈنلی اف رعلی ول یلم کےارشاداخرکی اک عمق می ہیں اکیتماردےددنیان 
عبت کے بھیشہرے کے لیے زیاددمناسب ہے۔(جائع تن کو ترالفزیٹ ۸٭ا مفا)_.. ٰ 
ین می راب ارہد ۱ ا 
حعفرت اما نلم بیترت امام شای حعخرت !ما احداو راک لا کےنزد یک ابق طسو حا سے پپیے دک لین از ٰ 
ہے خواومنسو را با تک اجازت دے پا نددے۔جقرتہ امام ما لک کے ہاں اپ مفسو لاح سے پیل کنا ای صورت می 
جات سے ج بک ا لک اجازت عاصل ہوا لک اجازت کے اشیردپکنا چا ئزیل ینان ایک ردایت کے مطا ای خرت انام ۱ 
اک کے ہاںمنسو کو یھنا الا لا نمور ے۔ ۱ 
اس ہارے می سنوی مل یی ہے کی اپتراودمناسب بجی ےکم رداپنی ملسو ود کی جا ےک یتر بکاراور مم کور گا 
ھی رٹ موم اس سکی مو یکو کرک رمطلو مو مات ف راپ مکررے۔ 
یا حکر نے وا لک یفضیلت ٹل اعاد یٹ 1 
(۱)حضرت عائکٹف بات ہی ںکیرسول اوڈرنے خر بایا اح میرک مخت ہے جوم رک مخت پش شمکرے ا کاب ےکوی 
یں او ریا اکر وا ل ۓےکیشہار یکن تب رم امتوں کے سا نی رکرو ںگاادرشس می استطاعت ہو دوٹیا کر نےاور 
جس می اسطاعت ن نزو وروز ےر کےا ل روز وا یہو کرد ےگا۔( تح این ماع ۲ء ال یٹ )٢‏ 
(۶) حطر ت سعیر ین ای شی او کت ہی سکم سے این ع اس نشی اللد ند نے ھا کیاکی شادی ہو (ییں ) 
پزانہوں نےفراا زا عکرلکیوںک راس امت کات نشم دو جم نک ال ذیاد میں - 
( ار لئ ر۷( 


او جج ارت کے 


نے جواب دانل 

















قیرضات رضره ۰_۵00 تشریحاتامدیںكت] 

)۳٣(‏ حفرت ابو ہربید یی اللرعن ہت ہی ںکرمیرے والد نے1 نپ لی العالی یلم سے تا پٹ کے پا باندکا×ھ 
اوران اے( سا ال تردیگ) ٠‏ الیم دی اور سے ا چھا اد بکھایا را ےآ زارکر کے اس ے نیا حکرلیا اس دہ ہر 
اب لگا اد جن ا لکتاب میس سے اپے می ہاور پہایان لا ئے ا سکویی دو جراٹو اب ےگا اور جوظلام اپنے ماگ 
اوراپے دا کا اد اکر ےت ا کا ڈناب ہے شی نے ال ےکہا اعد رٹ مفخت می سفر در ری تکلیف اٹھاۓ لیر 
نے چا پل زنانے بی ال ےک نمو نکی حعدبیٹ کے لے مد ین کک سخرکر تج :اوک رک می کہا وشن سے ددایت 
ہےدہابوبردوسے وہ اپے والد سے اورو ہآ حضبر ت لعل لی یلم سے روا تکرتے ہی ںک او یک1 زاوکردیا اود گرا ے ہم 
ھیادے ]کی بفاری ۳ع:۵ھ) ٰ 

(۴ )رت ئن ما فریاتت ہی کی سول اڈ نے را ددع تکرنے دالوں ام عبت بڑھانے ) بج بھی 
یز کی ملح این ما برع ۲ءرلم الد یٹ:٣)‏ 


(۵)حضرتعبد ای نعمرد سے ردایت ہج ےکی سو لال نے فر میا ادنا شع اٹھانے (اوراستعا لکر نے ) اچ ےاور ۱ 


تی کگورت سے بڑ ھک رفضیلت وا یکوئی چزتا ردنا فیس ہے۔( مغ این مار ج ٢‏ ء لال یٹء۱۱) 


() معرت تل بن بیاررشی اشن سے ردایت ہک رایکنن دسول الف لی ال علیہ وآ لم کے پا آ یااد کن کیا 


پاسول ا٥ی‏ ال علیہ ول لم بے ایک ور ت لی ہے جوخواصسور بھی ہےاو رخ ندال چھیان اس کےاولا نیس ہوتی ف کیاٹیل 
۰ اکی سے شاد یک رکا ہوں؟1 پل اشعی دآ ك نے زم انی پجردددوسرکی مر بآ 72 پم٥لی‏ الط علیہ وآ لرویلمنے پر 
ادیا رت یرک مب آا2 آ پیل ال علیہ دآلہ دم نے فرماپااکیائدرت سے نیا کرو جوشو ہر سے محب تکرنے دای ہواور ٠‏ 
خوب چتے نے دای پوکیوگیکھا ری اکٹ تی راکیب سابقہ امتول کے ما یہ تھ رکرو گال( سطن اپودا در ۲ء(۷۸۵۷) 
( )رت الوایوب سے ددایت ہ ےک دوفر ماتے ہی سک رسول ایی الش علیہ و ۳م نےف رمیا ار زی ایا ءکی 
سلوں یس سے ہیں ء یا ءکرنا :رگا امس وا فکرناءاو ربا کرنا۔اس باب می تر ت ٹن مل ان این مسحودہ جا نکش دکبدائڈ 
نار جا بر اود عکاف ےگ ردایت ہی عحد بیث اپ الو ب کن خر یب ہے۔( جا ت مرھد یٹ ۸۰ك۰٠)‏ 
(۸)مطرت اب ومزی اشعری ری الد تال ی خرے روایت ہ ےکمرسول اللہ صالل توائی علیہ لم نے ارشادفرایا: 
شن اشفائ سکود ناڈ اب متا ے ۔ پہلادوہن رجش نے الد تعائی ادراپےآ قا کا اداکیا ہو اسودوگناڈ اب متا ہے ۔دوسرا 
وہ شاک پای سن دگیل نکی ۔ چا نے اس اچیط رع اد بکھیا .رای نے ا یکنج اور تال یکی رضا 
یلزا کے اپن فا یش نلیا ۔ا لکیھی د وکنا اب تا ہے ۔تسراو ہف کہا کاب تا کچ رای نےش ر1 نکریی مکو 
ھکال ی لیمیا وراس ران لےآ یف کو کاراب ات ے۔ 
(الحامع [ادرمذیء باب ما جاء فی فضل عتی الا وتزویجھا ۔الحامع الصحیح للبخاریء باب تعلیم 





فیوضات رضویه (مرث) ٰ 
الرجل امتہ و اعله ؛المسند لاحمد ین حتبل ؛الصتحیح لابی عوانة ء شرجالسنة للیغویء المعحم الصغیر للطبرانی 
لصفسیر لاین کئیں“ التفسیر للطبریء التفسیر للقرطٰبی؛ الترغیب والترھیب للمنڈری؛ الدر المنٹور للسبوطی؛ کی 
العمالللستی -_ 
ا شرکمرنے وا ےکی وحی یں احاویٹ 
حیت نس بن میس فرس ظط کےگھ میس نین 1 دئ یآ وت 
عال و چھےآ ےجب لن سے بیا نک اگ تھانہوں نے1 پکی عیادت بہ تک خی لکرتے ہد ےکہاک ہہ مآ پک بر کل 
رز کرت ہیں1 پ کے اگل چپ کنا ونب محاف ہو مگئے ہیں :ایک ےکہاشیں رام تگلرنرآذزپڑ جاک و گا ء دوس رے ٹن ےکا 
یس پمیشرروز ورکھوں گا ہج سرے ت ےہا اکا حننی کرو لگا اورعوزت سے ہبیش ا نک رہو ںگاء اس کے بعد سوئی انیل ال 
علی یلان کے پا تشرریف لا اورفما ایا لوکویں نے یوں یو سک ہے؟ الل رکم ای الڈدتعالی ےنارگ بنہمت بہت 
زیادەوڈرے والا اورخو فکھاۓ والا ہیںء “پچ رروز و رکھتا ہوں اوراؤنا شی اکرتا وں نما زپڑھتاہوں اوروتا گی وں ہاور ماتھ 
سماتھوکوروں ےکا پھ کرت ہوں زیادریھوجومیری سنت سے روکردا یکر ےگاءدومیر ےط ربق پڑیں۔ 
مہ ۱ ' 
۱ 
ِ 





حرج اون جس دای تکرتے ہیں ارہ سی ال علیہ یلم نے ارشافمایا ہت نیا کی رت رھ کے باوجود 
نا کر ےد ہہ میش یں ہے۔(سطن داری :جلددوم:حد نہر 28 مدیٹمفع) 

حعفرت عا ئک شی او رخنہابیا نکر نی ہیں نی اکر می ال علیہ: نے پردزنرگ یک دانے سے کیاے۔ 

(نض داری :جلردوم :عد یٹلم 32ء حدیٹم9ع) 
شیا ک تق پچحض برا ہب اورابل مخرب کے اوکار 

آ ‏ ات الا لیا اپ افو کا ا ا ول نے شا فا تا ہاور شا سے اظا ہکا 
ٹن اہب کٹ لوگوں نے ر ہباشیت کے ٹن ری سپٹ سکرشاد یکوردحالپی ادا اتی تر تی یل یارکاوٹ مانا ےت در اور 
مضمیاس ا( یی شادبی شکرنے ) کواہم ای ہے ای ط رح دوعای واخلاقی تر تی کیل انسالی خھاہشات مٹاتے اورفطری جز بات 
د ان ےیضردری قراردیا ہے۔ ان لوکین کےنظریات داؤکار تصرف فطرت اسالیٰ کے خلاف یں پگ ظام قدرت کےبھی غلاف 
یی۔ 
" ر پباشی تک تقسور1 پکوعیائیوں می بھی نآ ےا اود ہندبوں می لپھی۔دنیاکے اودیی خراجب ہیں جیسے بریو مت مین 
دہ ای نزک “ادتقا ےد ادگ پ ساس انار 


















[ فیں ضات رضویه (جلمم) 
ےان ٹراپ مال شک تھردکی خرکی ہے۔شاد او کے بن نکو راہب کے لک روعائی ترقی کے لے رکاوٹ ۱ 
تراردپے یں مردبد اعحادت دوفول کے لے گھردکی زندک یکوان کے ہاں روحاضی ت کا ایل دا رف عقام دیا جا ا ے کا ںحکرنے 
رائےالن ن اہب کے ند یک ان کے مھا ہیی دوس ے دیج کے شی ( 0112009 ۹٥۸٥ا‏ ۹0۰07۹)شارہدتے یں 
چیک شادگ اش پاکرافھوں نے اہی حقیتگرارؤے۔ 
چنا نین لوکوں نے شادٹ یکر ےکوفام اق ادا ےاورگورت سے دورد ےکادریں دیا ہے اوردوعاٹی تی کے لے ای اکرنا 
_گزر جانا ےآ خرکاد وی لوگ انسائنی خواہشات اورفطریی جز بات سے مخلوب وک رطرج طر کی شی خرایوں اور اظاقٴ 
رائیول کے مب ہوئے یش کفطرت :کک خلا فکامو کک می مو ہوئے ہی اود برے ضر داہن حالات سے 
ناظاد : : 
ایر حر حاض می۲ اض ایل مخرب اورمخربزدولوگوں ن بھی شا کخیرا ہم تا سے اذرشاد سے انار 
کردا ہے۔ ان کے بے ہودونظ ریا ت کے ہمطابق انان ہرک یآ زادی کان رکتا سے اوداے ابے فْطر'بذبا جیما 
چا دیاوداکر نے ۱تیا حاصلی ہے۔با مالہمش انس نک اض مارک ٹوک ای ط رع شاد شس یکو ایند ادنگ نکا 
ای ہے :ان کے ہاں شاد یکا تقصور ےچھی تا کا مقعبدصرفٹنی خواجشاتکا ہو راک رن رنگ دلیاں منا نا مو جع مست یک رن 
اور تفر حکرنا برای ک مقررد وقت اور رث: کے لعذایک دوسرے ے چدا +جانا ہے مغ اماک کےلو کتصو را اوران 
ماش قد مب 2 والے ریا کے دگ رما لک کے افرادیھ وب مرد کے لج عورت دوست او رکورت کے لئے مرددوست 80۷) 
)٣٣ 04 ۰‏ نفظرے کےقت بے حیائی ےکی کے شکار ہیں۔ واضن محنو ق٣‏ تکاحیدے بےیاءرییٹرم 
وزارت ہیں ٹا کک مض قرف اوکمفل لوگ اخلاق وزٹموں اور ہودوٹٰ ور مو ںی 
داش کی خا رجا دینے اوران سی ےکی ظا ضباق ادل کک خلافت رکف بھ اکرتے ہیں۔ابلی مقرب او قرب زد 
لک نے اد لکوایککھیل تا شہناکررکو دا جم سک وع ےمفی ما ئک م شک رکرستقکاتصونح نتم وکیا ہے۔ نمانران اور 
اقار ب کا نام فنشتان مث گیاے- مال پاپ ادرگول کے درمیا نکو گن تائنہیں روگیا ہے۔ا ںین صورت مال ے خور 
ماما نک کے ید واو ریو لوگ بہت پر ان ہیں اوزور لک رکرر ہے می سک سط رح الن تاکن عالا ت اورانا نیت سو یاول 
تال ایا جا اورسوسا ماکان برائول اورٹرابیول ‏ ۓتفوظا رھ ہاۓ _ 
اح کےذد یئ خو ان پراسلام کے اسانات 
اسلام سے یں کے تقوق پامال تھ نا نکی جا نکیکوئی قتتحی نیعست دنت چک قرتی۔ دی ںککرئی 
تداونقرریقيی سال لیے جبکوئی مردچا ہنا اوج کور تکو چا اور رر چپاجتا اپ نا یش لن ےآ ا اوران کے ساتھ 
گی ملک روا رکا جھ جانوروں کیا جاا ہے تم مب رایک پچ بحور تک حکیت اورساراسانذابان لاقانوّی 
تھے 








سىۓےمج 


فیوضات رضویه (بل) (ہ4 تشریحات مدایہ ٣‏ 
ک یقت ہش ہرو ںکی کی ت راد پا ت تھا ا یکا لم کیٹ ہ رک مر نے کے بعدسو لی مائوں می بھی درا تکا اون رارکت 
کرمرنے والوں کے داوس می ایک ا لکیظ حا کی پھ یکل می سآ تیتتی .دای سب سے پیل ضورقم لی نل 
اشتال میم نے عورتوں کےےتقوق قائم سے اورعور تک نی تکوا ھا رااورق رآ کر کے النفاط بی اعلان ترما کہ 

ولھن مثل الذی علیھم بالمعروف (البقرہ ء۲۲۸) 

نی جی ےق ق مردوں کےگورقوں پہ ہیں دی جیئوروں کےتقوقی مردوں ہہ ہیں۔اسلام ےک مور تک تزلیل نت ری 
ایک وجال ای بے چا دای لیے تضورا ینیل ا غ تل علیہ یلم نے ور کی لی عال تکیھی ام مکیااودا کیے 
اصول ئن کے ۱ ۱ 

1) اہے وراشت شی حصدار ہنا بااداپے پاپ بھائی خاوند بے دخیرہ و کے مال تر کاو چا ئیراومطقولہ وط تقو لہ می کور 
کے یمن ررفرماۓ ۔2 جے سے نے والا سامان جن ا نک یککیستقر اردیا۔ 3 اے اپقی الاک دو چاحیداد یہ ملا یق د کرای 
می تر فکاعقی دیا۔ 4اپ ےن مرپراسے پورالودااخقیا رما 

اور ال رع نیدی ثیت سے گور تکومرد کے مساوئیکردیااورالن نر ای ےکور کو تی ے کا لک بلنعدکی عطافر بی 
اریم مل ا ےم زدکاش ری ککاراورد فیقحیات منادیا۔ 

خر چون اح ش لوت اسلا مر مردوکورت کے اشن ایک شرگیقی بی اداد ہی اغظا ط ہے۔اس لیے اسلام 
نے لاح کے اصول بقواحدمرر سے امیاں جیوئی ک ےق ق ضین سے تا وف ری ک توق پامای نرک کے ما 

(۱) اییاب وقبو لوا کال زئی حصہقراردیا۔( ۴٣‏ )مم ا دوگوا ہو ںکی مو جودی ضروریتھبرائ یی ۔( ٣‏ )عورقا کی دو 
می کی لی ایک ودشن سے اح علالی ہے ادردوس ری د وشن سے کا ترام ہے( عورت عا لہ اہول اسے اپن نا 
کاافیاردیمگیاادد نا اش ی کی حااتف یی اس پراس کے وٹ یکواخقارہنشا گیا 5 پیا کو برصورت ےم لکر ن ےکی ےکفوکالاج 
کیا۔ امرب ہنا مہ ایک محیدرلم مقر کی اددااس پرگودتکوپداپورااخقیاردیا۔ 7ش لیت نے دو صدو وق کی جس سے 
رش ہراشورت پرکوگی یس رہتا۔ غورتز ںکیچھوڑن ےکی ےقو این شع سے گے جنیں طلا تی اور عکہا چا ہے۔ 9 عور کا 
نان فرش ہر پر لازمتراردیا۔10ز ماشہ جاطیت کے درم ددواع کے برخلاف مر دو انی کعورت سے کا اعم دیاء اور پوت 
ضرورت :جو شرطوں ہے مش روط بت پابند وی کے سا ایک سے زیادہکی ا جات دگا۔ 


جال کی حدم أتی مان 


انمان با ہونے کے بعد جوا نکہلاتا ےئن جوائی کی یح کا ںگک ے۔؟ اس شی اخلاف ہے چنا ہرادا شافق سے 


خزد یک جوا یکی یی بی ںکی مرک ہے جیما چم ابوعطیفبیفر بات ہی ںک اک انسان چا مر ککاھرنک جوا نکہلا نے کا 
تی رتا ے۔ : : 














فیوضات رضویه (جلیڈ) 7 
تل اتقیارکرنے میں فقہشاٹی ہش کایان ۱ 
حرت سعد بن ال ئل ککتے ہی ںکہرسو لک رم صلی ال علی یلم نے حفرت عثان من مع نکیل (]نی میا نزک 
کے) سے کرد یا تھا7 تحضر تل الشعلی ئل ما نکچ لک اجازت دےد ےت پھ نشی ہوجاتے (بفارکا سم ) 
تل ک ےعنی ہی ںورقوں سے انتا ئ اورنرک ثائ ,نا ری ہضر تی علی السلام کین کے ہا نل ایک اپچھااور 
پبررضگل ےکیونلان کےنۃدیک دیداد یک1 خی عد بد ےک انا نگرل سے انا بکرے اورکا دخی رہ ہے یڑ 
کرے یلین نس طررح عیساعیت یا تن دوسرے خراہب میں ہکا اگنر فکردینااورلذائذ زظدگی سےکناروکش ہو جانا عیادت 
انی کی7 خر ع ھا جانا ہے ا رر کیکوئ بات اسلا مم ٹین سے پیش ریت اسلامیہنے حا غکواضسالی نگ کے 
لئ ایک ضردرت قرار در ےکر ال کی ابحی تکو وم کیاہے اور تایا ےکرلذائذ زندگی ےگس لکنا ہی اورخودساخت لیف 
برداشتکرن عیاد ٹل ہے گید ہبامیت ہے جھے اس دب فطرت می وکیا عاص یں ہے 
حضرت امام شا اتا ضرورکیت ہی ںکراف با زندگ زار نل ہکن ام شا یکا قو لگا نا کے بادے مل 
شریت اسلامیہ کے فیا مخاء کے منا شش کیک او لا کل مرف اتضلن سے ہے اورددسرے پک فلت 
پفس و یت کرنے باتکرنے) کے ارے میس ہے پنصرف صلی ملعبادۃ (عادت کے لے جرد بنا کے 


کیظرسے ے۔ ۱ 
جفت امام ان یکا مقص دصرف بیظاہر/: ےک عبادات میں شفول د ہنا نکارغا ی فو لیے اض سے ۔ اناگل 

تی نے م رجات می امام شاک بی ںاخ لکرنے کے ہو ردام سی بہت یلیکا ہشن سے بیابت بدجاتا 
ےکر دیفی رواب ر نے کے مقا ریش تاب مار کرای اأفلے۔ 
۱ پہرکین حطرتعان بن مضعون نے جب ضر صلی اش علیہ یمیعن کی اجازت چا ئآ پل العلی لم 
نے ا کی احجازت دی سے انارک دیا کا سلرانوں کے ہاں شا کے ذر لی رافزا فی لکو ین دکرتا تھا 
کےزرلجددیا ے3 دوشدا سیتقق ج لیو مو جود ہیں اودد می شکفرد اٹل کےخلاف چارکرتے رہیں۔ائی سلسلہ 
: 27 سے راری رت سعد نال دای نے سیکا صلی او ولس حفرتعثا نیت لک ابازت دے 
یتال رب اپ پیر لم یہی عورق ںی ضرورتن پل ہیں حور قوں کت علق سی رئیش جا 


ِ ہو کاخوف رہتا۔ 7 و کی ےکآ ضر صلی دحل لم حضرتعنا نکد 


سسجہےے 











فیوضات رضویه (لاثم). 
عٹی کا بات ند یئل امام ا لدا رای خ تکوش کر ہے ت ےکی کان کی ماخند ہو جاے ا 
ححخفرت سح دکی مرا دیزی ہو جا ای تم یوک ینمی ا1 آپ کیٹ یک ڈاتاجالتیںے۔ -' 
اورعلا ٹوو یکچ یں یقرت سعدنے یہ بات اوج ےآ اکا نکاگان پیٹ انگا+وجانایا ات ہے ھا اگل ٹایگان 
تقیقت وواقہ کے خلا ف تا یھی ہو جانا انان کے بے مام ہے نوا وٹ عمرکا ہیا بی گ رکا ال م وپ جانوروں ے 
بارے ش جان لینا چا ہی کہ برا چان رگ یکر عرام جنیر اکول لج کھایاضہ جا تا ہواور جھ جانورکھاا جانا ہے ا کون یک : 
چون مم از اھ ےکن بد رہ رام ہے انوہ ںوھ یکرنے کے پارے میں ذکوہ ہلال علامیودیطائق نے : 
کی ہے بک فقنٹی ا یکتاہوں اوردرفتاراود ہرال یش بڑئیعمراوچھوئی مر ایل سے قرف کا کیاکی 
کنا جاگڑے۔ 
یجاب :قول کےاج ام کابیان : 
الیکا بعد بالايْجَاب وَالْكبُول بلفکبر تَا عَْ المَاضیٰ) 7 القفَهرَان . 
۱ انت للاخبارِ وَضعَاکقذ مجلٹ اانشَاء شَرْعًا فَلْقَالِلْعَاََة ۔ 









تیر : 
خی اعاب دقول کے دا یےافط سے ذرےہنتدر مان دفو ںکامی وپ بی ےکک کیہ 
اف ماضی کا گر خاز کے لے ایام رگا تارے بین وکے لیے ما یگیاہے تک یشردرتکرہدا 
کیاجاۓے۔ 1 
نیا ںکیله ین ما یکوشتی نکرنےکابیان 
لامک بدا دم نئآ دی لالح ھت ہی ںکرمنف نے می داش تتت یکا کے ماش کے م ےک تا 
پلو رش کے ہوٹی ہے ۔ ا لک دلل یہ ےک مفارغ کے می کا٠‏ اکن نکیا جا ےتا می حال ادا تال دوفوں زبانوں ۷ا 
احائل ہے۔لہااخا لک وجرے دوسا ہوگیا ٹیس بای ما یکا صیضہد گیا جم سکومصنف نے اغقیا رکرلیاے_ا اکر چا کتھیر 
اخبارکیل ہے لیکن دلالتصربجھڑگی ای ےق ہے بش الاض کاب الگا ا یرت ) 

سے اق رارحا کے عدم اعتبارکابیان : 
۱ لی رج تی نے ابق کتاب می ذکرکیاہ ےکی مرددشورت می لہا یں ہے اب ال نے بل تقای ھا ۷ 
اقرارکرلیا قاس اقرار ے میا نہ ہوگا کیوکہاتقر ار حابت شدہ زی خجر ول ہے چ ناراد ےک ا نکا شا یں تس 


رح خر یوق یش ت کا معابلہ ےکر دوفرلیقوں نے بن کااقرارکیا عالاکہ لئ شی اس اقرارے بیع مضعق رن ہوگی۔ 
ہے 


















[فیرضات رضریه (لمث) 


ال یش نرلور ہ ےکم دوکورت ے“ اہول کےسسائۓ براقا ارفاری می لکیاکہ''ہم ہیوک اود ہیں "اس سےا 
معن ہوگا۔ ای ط راگ رد نے ار ارت کے ہار ےم لکاکہ یی رک نی ہے اور لکوذت ن ےگ کہ کہ ران ے 
زس ےنا ضعتقدن دگا۔( ما وی خرن اج ۱۹ء دی ) ٰ 
علا مین ند سمعان یت کلت ہں_ ۱ : 
مردفگورت ٹ ےگواہوں کے سسات ےک اکم مدکی خاوخ ہی تو شیائح ن ہدک می ختار ہے کین فا اشا ت کا٢‏ م سے اور 
اقراراشا یش وت گسانہار ہوتا ہے بجی وجرہ ےک اگ کی نے کی دوس رےکے لیے اپنے ما لکا موا اق ا رکیا تق دبسرے کے 
لی ےککیت بابت نوگی و غ تی لام ) الیم رد کیاگورت ک ےتا قکہاریر؟ ریا وکیا ہے اورگودت ت ےکہابرمیراخاوند 
ہے گال کے سسانئے ال اتقرار سے اواح نو٤‏ ایک اقرار پیل ےم جد جن کے بارے می خمرہولی ہے تہ یہاں نا 
موجوڈیں ہے۔(ححائة المفتین کاب النگا:۰۱١ع)‏ 
اییاب و قول اوران کےک ہن ےکی شرا>اکایان ٠‏ ۱ ۱ 
کا ایجاب رقول کے ذریی نتر ہوتا ہے اوراییباب وقبول دوفوں ماضی کے لفظہ کے ساتھ ہونے پاٹ (لن ایائز 
اتا کیا جات جس سے یبا تنگ جا ےک ہلا ہ چلاے ) ی ارت لو کہم نے اپآ پکقہاری ز وی - 
ٰ داوس تکادکیہمردسے ہی کرٹ نے فلا ئودتکاج کا نام ىہ ہے ہار ے اذیا کیا اراس کے جوا می 
. مدکی نے موک یجاب یل ےگل ایک اشک کے ساتھ ہہ تکورت ی کک ہبج ے ٹیا حکراو اکور 
کاو :مردے ہی کی ےکرٹلا لاقودت ےئ کانا می ٹا کراواوداکی کے جواب مر مردیہ یکر نے ہکا ںکرلیا۔ ال 
کا دیس ہو یے مردی کک کی نےتہا رےماتھاپنا ا نک رلاا ودای کے جوا کرت کی کہ متظورکرتقی ہوں اور 
مر درگورت نے ال کک کرک یاغم نے اپنےآ پکیرئیزو یت مل دہا؟ وہ 
اس کرک باقع نے ےق لکیاادوداکی کے جواب می ںاکورٹ ( ال شر نے دیاباہاں می نے قو لکیا کی ےکی ہجاۓ ) 
مرف بک کہ ا دیا۔ یا ہاں قو لکیا( لین لفز×س نکی تذل صورت ٠‏ لگ کا ہد جاتا ہے۔ الہ تگواہوں نے 
امرف یکن ےک ہام ہوک نخاوند ہیں ءفیاں کی ہوتاں 
سد خر ما یجاب ول خی اض کائفذاستعا یکر ضردری ہے ایر بی ضر دی کر ایچاب ,قول ما کر 
ودنٹ یکالفظ استعا کیا جاۓے مل یو ںکہا جا ےکم نےتھارےسات نا کیا تہادرے ساتحدقے دہ کیا یا فا 
ود کے مکی دو الف استدا کیا پا مالی ںکہاہا ۓ کش نےتمہاارےساتھنکا عکیایاتھاارے ساتھھ تو کیا 
ا راد کے مع یکوکی دوس الخط ا تما لکیا جا ے_ 
گا مفلپ سادا اکر یی مردلوں سکیل ٹیا وگ الو کیج تہاراشبرمرگیپایں 
سے مم خ. 











فیوضات رضویه كم) 
مم یی ہیں ۔او رفا دا کاپ نمی وص را طۂاستوال کیا جا پیککياظطا تا لکیاجاۓ جس 2 
کی اکا مفبی مھا جا ا وت یی چائتز ہے بشرطیک ولفط ایا ہویٹس کے ذ ریہ ےکس ذات کا لک کی تل ایال حاص لک 
لیے اط اص قاط تمل ای شا ای دک نوں یکر نےابك یت کی کرد 
ا نے اپ اتیل بلدرصدقہ دید ا ن تھی اپ ات کا لک بنا داالوں سی ےکم ےکی ا تر 
رپ شش یدلیا درا سب کے باب مردی سکم نے قد لکیابشکن اس کے ہدن ےکا ایک ٹر یگ جک 
کلسم نے اس لفظ سے مکاح مرادلیا ہواورکوئی تاس پر دلال کرت ہواو اگ رکوئی ریت ہو قول کر یوالے نے شک کی مرال 


تقمدپ کرد ہونی گواہوں ن ےچ ولا وکا نفط سے مراداحع خواوانہوں نے می قرید سے مھا اتا دینے ےھ “ 


کے 

اییاب ول کے وقت عاقرین ( دواا دن ) یش سے جرایک کے لے دوسر ےکا کلام خنا ضروری ہے خواووہ 
بالاصالة( یی خود) سن خواوال کالةز من ان کے وکیل شی ) اورخواہ بالو لایة سی شی ا نکاولی سۓ ) 

ایجاب وقول کے وقت دوواہو ںکی موجودگی ناک ہو ےک شرف ہے اور وا دخواہ دومرد ہول پیا ایگ مرداوردوگورٹش 
ہوہگواہنو ںکا آ زادہون ضروری سے لو یبا غلامگواہو ںکیگوای ممریس ہوگی ای طر حکواہو کک حا اورمسلران ہنی 
ضردری سے سلرا و ںکیگوادی رحال می کال ہگ خواو و پروی زگ ہوں نا فاسق ہوں ادرخواوان پر دتف اائی جا گی بء- 
مگواہو ںکا نا ہونایاز وشی نکا رش دارن ہوناش مل ے٠‏ 
شہادنت اح شین ناجنا ومعزورو ںکااخقبار ۱ 

چنا ضرا نعل کوابی اورز وشن کے رش دارو ںک یگواہی مع گی خواودہز وشن کے یاان یش ےکی ایک کے بی 
کیوں شرہوں ؛گواہوں کے لے ضروری ےک روہ ووٹوں ایجاب وقول کے الف طکولیک اتی اوسر لی لک ہکا 77 
: ہےکوان الفاط نی بھی ( ملا ایجیاب وقو لی ایی زبان شش ہو سے دہ ضدجاتے ہول ) اگردوٹو ںگواہ ایاپ ول 
کے الفاظط ایک ساتھضیل پکی رگ :ئک ضس ما نیس ہوگا۔ اکر نٹ نے سیا دسر ٹس س ےکہا کی رظان بل 
لڑ یک ہا ظارنش کے۔ ا ہک ذواوراہ نل نے ام لٹ یکا کا ا باپ او ایک ددسر۔ ےمردکی مو جودگی می کیا تی جات 
ایک نگ راپ موجہ وق پھردوں مردوں ای مر داد عو ںکی و جودکی ےشکا درس تو گا 

:. یہاں ایک سوا لکیا جاسکتا :اح اق انھا سے ہے تی یک ای جج ےیل کےثابت ہوگیا لیکن ایس کے 
لئے تی ؤک رک یکئی ےک مہ اضف کے می سے زر یی تقد وکا ہے بی ماضی' اخ کامضوما دا نے کے لیے وش ےک کیا 
لئ اےالفظ اتا لک/:اچا سج جواشا رکفو یرد لاک تکرتابھ- 
۱ سپٹ ط ا ے شی طوی انا کام ندم دیاگیاہے۔ اکم وی انقیار سی 
کرحتم 


وپ 


اس کا جواب انہوں نے دیاے ضرورت 














ےڈ داے۔ ۱ ٍ 
یہاں مصنف نے جوافط'” مامتا لکیا ےس سے مال ام ہے .اکر نف نے اس با تکاعراضت 
ٹپ کین سیاقی بات ای بات پ دا کرت ہ ےک ایاب کے ل نل ام کا ینہ استعال ہوگااورقول کے اتل ماض یکا 
مزاتمال ہوگا۔ ۱ 
أآ ویش کے ند یک الفا ظثا ںکانتی میان ٠‏ 
.مروف شض مل رکیکھتاہے۔ (۱)ابراتیالا وجب وکا میک ۸ یجس پڈ پا جائے اوراگرخودمرداورگورت 
کر لم مین پڈ دس وں ربز ان کے علا کی اور بان ہش بی کت ہیں مض ردری ہکا الفا ہیں جھ 
لزغ نو یٹ “کے ای اکرچات تب یب ےکا یی کال امیس ال 
گی 1 ۱ ِ 
)6( ھراوورت پان کے وکیل جوصیضہ پا ہے ہوں انتا کاتصد رکچ ہوں یئ اگر شر دم داد کورتمیغ پڑوزے 
ہل گور تکا "رك فی کن ا تصدرت ہوکیدوخو وا مردکی یو تر اردےاورم 1قٹ از یم "کنا 
قمدے وکنا کاپ گناو لکرےاداگرم اوت کہ میفہ پور ہوںۃ ا ے'اور 
ك٣‏ کے سےا نکاقصد ہی دو ددرت جنبوں نے شس کل یا اک دصرے کےمیاں ون جامیں۔ 
)۴) شی عیہ و و کا ای ہداضردرگ اور با ہل نانتا رک ہواگرودول ان اس 


گا جات کےانیرا نے لے میفہ پو ملا ی اٹل ہے اہن لک اجازت کےساتوکگ م اٹیل ہے۔ یں ہاگرسی ہ6 ٠‏ 


ول گرب پڑ ار ا کا مرح ج۔) اگنود اور کول او صیغہ پٹ دہ ہو تونق کے دتتگورت اورمرد 
نکی لان کے نام لی یا ان کا طرف اشارہکریں۔ بل ج نٹ سک یکا لوکیاں ہو اکر ووکسی مر سے 
کے خدی بجی میم نے اپ یو ای تار کاو رد "گیٹ "شی قو لیا 
کر دتتا روش نأ سکیاگیاہذ مق ٹل ے۔(+اہنیہ.٭ عاام) 
(َحَية فی ور میم عئ اتی وبِلاکر عن نعل بن انز 
زی فَكزَ رك دا تل بالیگاج وَالوَاجۂ بَرلی ری اح 
لی ا هن شَاءَ الله تََالی ۔ مل 
اھ 


سسے 








فیوضات:رضویھ (یلتم) 
اورشکاح دواے الفاظط کے ذر یھی مسعتقرہو جا ا ہے جن میس سے ای ککیتیرباصھی ےکک ہواود دوس ۔ ےکا 
سے ی ےکوئ یفخ بی کی : غم میرے ساتجحد اد یکر وعورت ے: نیس نے تہارے ساتھشاد یک 909/۳ 
یا مین کی کر نے کے تارف بوگا سیت اک وہس دو طرف سے دل بن کنا ے جیا ایی مقر بائل مز 
کوبیا نکر سی گے اع شاءاشر . 
یجاب وقیول کےسیغوں سےافعقا دنا کابیان: 
علامعلا ؤال من بی ات علی ال ح ہک ؤں۔- 
اعیاب دٹولی می ماش کال ون قردری ہے دظف لو کی نے ایا با کا مک تھے فا غکیایا و 
تبرے نکائ میں دیاء دو کیٹ نے اپنے لی یااپے بی ما کل کے لق لکیایا ایک طرف سے ام رکا صیض ہو دوس رک رف 
سے ماش یکا ءعلا یو ںک رب جھدے اپنا نیا ںکردے بات می ری اکورت ہوجاہ لن کاٹس نے قبو لکیایازوجحیت نل دیا ہو جاۓےگا 
ایک عطرف سے حا کاعیفہہ۔ دوس ری طرف سے پاضیکاءضلا پٹ مھ ےابنا لگا حکر نی ےا لن ےکہاکیا تق دکیایای ںکہ 
یش تو سے یا نکرا ہو ںآ ن کا نے قو کیا تق ہو جا ۓےگاء ان دوٰوںفصورقوں یش پیش کول کی ضر در تم لک 
سے میس نےقجو لگیا۔ او راک کہا و نے اپٹ یلک یکا ججھ نے کا کرد یس ن ےکا ارد کک پا ہین یہک 
میس نے تو لکیا ثا شہہوگااودرآن ففھوں ےک یا عکزوںگایاقجو لکرو ںگا ڈیا نیس ہوا ٠ ٠‏ 
(درمارہ ع یل ۸م تاب النکاح) 
علامیی بن گرز ید تق علی الع کھتاؤں۔ - ۱ ۱ 
مض ای صو رش بھی ہیں جن مس ایک ہی اف ے یا ہو جائے :لا پا کی بلک ےکا کرناچابتا ہے اورول 
بجی ہےتذدوکواہوں کےسا نے ات کید بنا کاٹی ہےکرشیش نے اس سے انا ا عکیا ال کال کی دوٹوں ناباغ ہیں اورایک دینش 
دوو کا ہے ہام ددکورت زوفوں تے اکٹ کوکی کیا۔ ا دک اویل نے یہک نے فلا کا فلاں کےس رات ٹیا کر 
دا ہوگیا۔ ان سب صودقوں میں قو لک یھ عاج نی (ج ہر دنر تاب الکاع) ‏ 
انتا وناب الفا شی کانتی بیان 
۱ ََنعَفَة ينَفط ایْگاح وزج روَد رَشِنِْ رس وَقَالَ الشَافسی 
رَحمَۂ حمَۂاللڈ لا َنمَیۂ ا نمو اگج والزرنھ لان التمَلِيْكَ لَیْسَ حر 








سک 


تا ا عنہِلنَ التر زع یں رَايِکاعِ ِلصٌّجء ولَاصَمٌ وَج بَينَالمَاِك 


وَالْمَنلْزْكَةَتَمْلا. 
کھتے..(إ(' ‏ یں 












١‏ فیوضبات رضویه (لمم) 
ڑے َ 






گاج وَالسيِيَكرِیق الْمَجاز ‏ : 
ڑم 
پ(ماع فیا ایز تملیں ادرمرر کے ذر یھی مضعق بد جات ہے لام نی علی لص فراتے ہیں نے 
صرف فا ارت ےذر دی معقدہوتا ہے کیک ولیک اس کے بارے می نی فوفس رکتاادراسے بای طور 
رگ اتاپ نکیا جات سا کی وی ےک نف تو مسغیسق(طانے )کے لے استال +رتا ےاوراتط حضم 
(دونے )کے لئ استوال ہوتا بے لکن ماک اد لوک کے درسیان نل کےاقارسےز دن ہو ےکا میں پاا اتا 
ری دحل ىیہ ہے : جب تمللیک' مک رق کے واسٹلے سے لک لہ کے اس کل میں جن کا سبب ےاارے 
ات نا۲ لگ غاب ت ہولی ہے اور سیت ما کے اخقبازسے ہی _ 
تملیک اتی ردانےالفاطے اذعقادنکا مل نذاہب ار ۱ 
علامہرالرن بج ری ککصت ہیں ۔فتہا وشواع ماللی اب ہکا معلہ پرانقاقی ہ ےکہاہلے الفاط ولیک کے 
1 لوم شقل ہوں ان سے عق رفا درس ینیل ہے رخ یدفروشت دصدقہ دخ ہیں 
شوائع دحابل ہا نے پریمی نف مو ںکہ ج بتک قد اہی ےالفاطنہوں جومصدرا نیا یا تج سےشتق ہیں 
۱ ارآ درست نہ ہوگا۔ یں 23 
ہا ما اف کے نز دک :جن افاط ے پیا مضعق جو جا تا صاحب پدایرنے انل با نگردیاہے۔ رش نکاحظ 
آپ ایک خبارت ٴ کر گے ہیں ۔( کاب اللقہ :اع بل ا۳ءاوقاف تاب ) 
٠‏ لف ہہ ےاذعقا دا یس نیٹ یکی وین لکا یا نا 
خر تل جن سح کت ہکایک دزہ کک ورت :سو لکرمی مکی علیہ یل مکی خدصت ‏ حاضرءوگی او سکنےگ کہ یا 
ہوالل(ص ال علیہ ےلم ) نے اپے کپ (ع ان علیہ بلم) کے لے ہدیا کہہکردوگودت دی گکھڑق 
دق یہاں کرک رت لی الف علیہ ڈلم نے ا کی بات ککوئی جواب ند باودابھی 1 پل ال عل ےلم خا مرش ہی ھک ایک٠‏ 
تمالکھٹرے ہو او رح ک کہ یارسولاںڈی٥لی‏ الل علیہ ول م1گرآ پ امن قور تک ضردر تنسو شرکرتے ہو تاس سے مرا 
: ا اکر ہے ۔آ پیل ال علی یلم نے ہو چھا کیاتتہادرے پا کوک انی چز ہے صقر نمور تکوم رش د ےسیو؟انہوں 
إ نے کیاکر توبن دک مل ددرت میں باند ھھ ہے ہوں میرے پاى کذگ اد یٹ ۔آ پسل یل علہ لم نے فرمایا چا 
آرلجرزمرژ: اک چردولد کی انگڑھی می ہو جب ضھالی نے بہت تا کیا ندرا کوک نی کی بج رآ مکی اشعلے ٠.‏ 














فیوضات رضویه (جلكم) 
نے ان سے ہو چھاک کات ہی ں 7ر7 نیش سے ھی دے؟ انہوں نے عوف شکیاکہ ال فلا فلا سو رتس یادژں ٠‏ پ 
ا علیہ یلم نے فرایاقرآن میس سے جب ہیں اد اس کے سب میں نے تہارا حا ا لگورت سےکردیاسادریک رر 
یش ببالفاط ہی ںک ہآ پملی لعل یلم نے فر مایا جائوٹش نےتمہارائکا ئا عورت سےگزدیا۔ اورایک ددایت ٹل بلاط بل 
کی پل ال علیہ نلم نےڈر مایا ویش نےتہارالکا ںا لکوذزت سےکردیا تم ا لکیق رآ نایم دیاکرو- 
۱ (بزاری لم کو شر یف:جلم:صدمڈٹبز 70 
نب کر یل ال علیہ یل مکی حیات بارکریش ریگ اک ارک عورت اپآ پک تحضرتتمل ال علی لم لے 
دی اور پیل ال علہ یلم اس کےہبکوقو لکر یت قرو ور ت؟ حضرتسلی ال علیہ یلم کے لے عطال ہو انی فارر 
پیل ال علیۂ یل برا کا در د ننس ہوتاتھا۔ یا سی کے لے :ہآ پل ای لم کے وقت میس جائ تھا اور اب 
پائ نے لآ لی وف لیم کے خداکس میں ے این صرف؟ پیل الف علیہ لمج کے لے جائتھاچن یق رآ 
کیا ہیاعت اس بد لال تل ے۔ ات 
: اوراگرکوئی موم نورت اپ ےآ پک وک رہل لعل لم کو کرد لئ م لین کے افر فا 1نا چاے) اد 
تب لی ال علیہ ؛للمچھی اس سے نا حکرن چا یں قد وگورت ال ے- ۱ 
بس ہارے م رفق تفضیل یہ کحرنت امام شالہی کے 2د یک خیرم رکےلفطا ہر کے ذربیہنکاح کا جوازصر فآ فضرت 
صلی ار علیہ لم کے لے تھا سی اور کے لے ایس ہے ج بک تی لف یرہ ےکلفظ ہی کے ذد موا کرات سی کا 
لئے ات سیگ روس صورت مغ کاذاجب نون صر فآ تل اڈ علیہ یلم کے لئے الہ اروگ عورت اپآ پک رکا 
منص کے لئ یکر اورو ٹس اس ہرکوقو لکر لےقو اس ہبہ کے ڈربرددفول کےدرمیان فا ںچٌ 7۳۲ ےگا اود نی 
مرٹل واجب ہوگا اکر رد گودتم کول کر نکر ے بام گند یکیوں نکر دےلای کک کے مطابی ولا آیت 
کےالفا ظط (حَفْصَهَلَلكَم 39۔7۷1 اب 50 :) کے عم می ںکیاپ ےآ پک وی۔کرد ین دالی گور تکا مہو اجب ہو ان 
علال ہوناصرفآ پیل ان علیہ یلم کے لے ہے۔ 
فا ظط فیا یی ل قرائ کا نی مین 
تج ظا لج ہار اف ےکی جمو موی ال یی کھت ہیں ۔جن سے فودتے کک یس7 چائی ے: لا بب: 
ماک :صدقہ رع بی بشراوگران می قریدکی شردرت ہےکگواوڈے ٹا یلیک نے دوسرے ‏ ےکہائش نے ابگاہہ 
ویڈی ےی 3 اکر جا چتا راع ےٹلا اہو ںکاباکرن ےسا ےکنا اک ذکر ور اخ وگیااہ 
اگرقریعہ نہ ونگ رتا ہے ٹیش نے جیا مراویا ا اور جے ہدک دو کات کرتاہے جم بگجگی فکاح ہے اور گر وتصد نہ 
بیالفاطظ سپا اع ا ہےست یدک عاجص تن گر جب ایی تین پایاجا 








: 0 0 ٍَٰ 


کر ےت بب قراددیا جا ۓگااودآ تراوقور تک یت 











فیرضات رضویه (لاثم) 
جس ےمعلوم ودنا کیاکی ق نیل لا معاواللہ مسیائورت سے زا کی درخھاس تکاءأس تن کہا نے اپے آپ 
تھے کر یا ءا ات ےکہا تقد لکیاق نیا تہ ہوایا ال کے باپ نےکہایلڑکی خدمت کے لے می نے تھے جبگردگی ای نے 
تقو لکیاق ناکرا افنڈ ےنا مراولا ہو جا ۓگا_ 

عورت س ےکہا نیرگ ہوک :ای تن کہا لن اٹ تی ہوک یرت ےکپاجونل ات کا می ری ئورت ہوا کی نے 
تقو لکیاائورت نے مردس ےگہائل نے تج ے انی شاد کی مردنے قو لکیایا سرد نے عورت ےکھائھ نے اپ ےکم رییعورت 
کیا ,سن ےکہاکیا نان سب دق ٹل پکا اہو جا ۓےگا جم کور تک بائن طلاقی دکی ہے سن ےگواہوں کے سا نٹ ےکہائیل 
نے اپ تر رف دائی کیا مردن ےق لکیا کا ہوگیا۔(عا نشرک ہاب الاب ) 
جن الفاط ے انعقادلا ںیل ہوتا ۱ 

تھا مال بن تا ءاحناف سک ےکی جوم کی حا گی کھت ہیں اب یٹ ن ےکی کاپنا می کے پا سپا ءان 
پغام لے جانے والوں نے وہالں جاک رکہاات نے اپنی یئ دگی ٠ن‏ ےکبادی ثکا نہہوا لڑ کے کے پا پ نے گواہوںے 
کہاء ٹیش نے انل کےکا نکا ظا ںکیل کی کے ساتقداپنے مہ کر دیاغ مگواہ ہو جا پچرلڑکی کے باپ ےکہاگیا کیا ای نل 
ہے؟ اکا ےکھاایائی ہے اورال کے سوا بج کہا مت ہہ ہ ےک ہکا کاتجد یدک جاے ۔لڑ کے کے باپ نے کی کے باپ 
کے پاس ام دیاء کان کہا نے تو ا لکافلاں س ےکر دیااہے ا ن ےکھای ‏ تذ اث ےکہا اگ ر بس نے أس سے مکاح نکیا 
بل تیرے بے سےگردیا این ےگہائی ن ےق لکیاہعدکسعلوم ہواک ام ڑکیا سی ےنیس ہواتھا اک ہوگیا 

او اگگورت نے مرد کہا نے تھے اپنا ا عکیا اش ما ہک بج ا 
یں مردنے قو لکیالو ا ہوگیااد مز تکوانقیارد اجب چاہے اپ نےکوطلاقی دے نے کا کل خیارردیت خیاریب خیار 
شرطمطلت یل ہوا مردکوغیار ہو یاکورت کے لیے یادوخوں کے لے .جن و نکاخیار ہو باک یا زائرکا ملا ان در ھے ملاع نہ ہونے 
اش ناک ا شر طک یک خوابصورت ہواوداس نک خلاف لا یا مردنے شرط لگا یک ہکنوارکی ہاور ہے اس کے خلا فیا ہو 
جا ےگا ا وط اط ۔ مو نیکورت نے شر ط گال یم زدشری وا عہائی ناک رکفو ہے نا ہوجا ۓےگااورکور کو ھداختیا ۳ل 
ال شرطپ رفا ہوا اکہ با پکواخار ا لیا ہوگیااوزا سے افتیا ایس( عا لی ری کاب النکاب ‏ نا ٢ء‏ روہ وت) 
نقزشانھی کےمیا الفاظ انعقا رثا دو یں 

امام خالقی کےنز ری لاح صرف دوالفاظط کے ذر یج منعترہوتا ہے۔ ایک کا ا درد ات6 ان مصفف نے ایل 
اتک دضاح گی ہے امام شانقی ید د نے ہیں :لف تھلیں فا کےمفپوم پر نب تق طور پر د لال کرت بےاوردی 
اک ود پر لال کرجا ہے۔ اہ لکی وجہ یہ ےک لفظقے وت کا مطلب ایک دوسرنے سے انا اور لفظا ٹا ح کا مطل شک رن ہے 










جب پچاکوں اپ گرطا تق دے 7 












فیورضات رضویه(۷ث) .۰۰ (ت4 
جن اک کول :مین یزوم پل ہوگا۔ 
اق دنگ رفا طلاگم 

یك بط اعم سخ لونمزد تی لمع لالط لام( 
فی الصَحیْح نَا لس بب لبلب لن( ک بلفظ طلاتعَةزَلاخلار 
لاعفا 2یہ کا بلط طالَْىيج4 لها تُرجبُ الْنْكَ مُضَکَاالی. 
ا بَقة الْمَرْت ۔ 


۰ . 


رم ٰ 
اورتکاب' لقاع کے ذزرنیکھی مضعقدہۃ جا ہے اور قول بھی ہے نکاس می موازکیصورت پائی جاتی ہے کال 
کے مطابقی می لخظ اجار کے ذر یج منعقنکیں ہوتا“ کیوک ہم کک مت کا سی نمی بن سا( ای ریغ ملف ابا تال 
ارہ کے ذر ہی بھی منحقڈیں ہوتا اوران کی دیل ددیا ہے جم چیہ یا نکر ہچ ہیں ۔ اور نہ فی لمظ دصیت کے ذر ہج نع 
خوتا ہے کانکہ گی تکا واج بکرثی ہے ین ا کاگھموت کے بھرننز ہاے ) 
لنطقےانماوؤاں۷نآقیض+م 

علا ا نودا با کی فی عل ال رح ہگ ہیں معنف نے کےا قو لک یا تا کےافط سے عق موجا تا ہے ۔ڑعق بے 
کرثورت ا فرح کم اپ ےآ پ یں دای لک پاپ کک ای نات ات می کے دی اورد دشرا کا 
ے خو ای رکرے او جواب می کوک نم سے اذ کا منعقدجو جاۓ ۔اما محر علیہ الم نے کاب العدود مس ابی طرف 
اشارہگیا ے-۔ ا 

مام رامش سےقول سے یچ کیل مصنف نے کا ےکونک اما نم کاتو ہک وکائ ب ک انا ےنت 
یں ہوتا ا نکی دحل یہ ےک ٹوا خائ لعکی تکا نام ہے بت تصرف ما لکی کت کابت ہوک ہے او ربا وا یکلیت 
لیس ہے چیک ہماری یل ہہ ےکر جود مال یناز کے ہے۔(خناپیٹراجداي ءا ۳۱۹۰۳ء رت ) 
لفظ اجار ےناج کے عم انتقا دکایان 

علامہانپنووالا ری ضقیعلی اکر گنت ہیں۔اس کے بعدمصنف نے یہ بات میا نکی لظ اجار ”کے زر ہیکھی 
ذیاح منوفڈیں ہوتا۔ا ار ہکا مطلب ہے ہکس یف سکومعاوضہ د ےکر اس سےاک یک خدمات حا لکر کلاس یرازم 
ا خردورکنا انل کے پارے میں مصنف نے می ففظ اتال کے ںی تقول کے مطابق مضمقیس ہوا شارکین نے پ 


پا کو ہے ١‏ 





























فیوضات رضویه (جلٹم) تشریحات ھدايه 
إت میا نک ہج یف نبا کے ند یک اس لف کےذر یھی وکا منعقدہو جات ےگا 

مر قولی کے قال مامگرٹی اوداشہوں نے ول کےطورپرق را نکی یآ یت یٹ کی بے ”تم یں ان ےاج 
رےرو۔ ً ہہ 

ا لآ یت شل اج سے مرادمہرہ اراس لخط کے ذر یج پارڈ فا مفہوم بای ار پا ہے لکن صاحب پداریامیہ بامتد 
با نکر تے میں :اجارہ یٹ لآ دی متقل کاىا الک نی ہوتااسس لے ا زی طوربراس کےذر یج فا کامطہوم با نکرناٹھیک 
یں ہوگا۔ائس کے بعدمصنف ن تین الا ظط بیان یئ ہیں- ۱ 

”اباحت''[فکوی چس کے لے مرا کرد یار''اعطال لکوت سی کے لے علا لکردیا۔'اعار کول 
چز یکوعار یت کے ( ماش ) طود پردنا۔معلف نے ہہ بات ا نکی ہے :ا لک وجردی ہے جم پیل میا نکر گے ٠‏ 
ہیں مصنف کےالن الفاظ سے م رادان کے ببالفاظ ہیں :یسب الفاظا لک مضہ کے لئ سب بکی می نی رکت ن 

ای کے بعد مصنف نے ہہ بات میا نکی ے :لفظط وحیت کے ذر یک اکا منعقڈییس ہوتا۔ یہاں سوا لکیاچا ' 
کن ہے :ج بکوگی نی کی دوسرےکووعی تکرتاہے نے جم ٹفش کے لے وھیص کی ہے دوس ما اما لک بن جاجا 
ہے تاس لفظط کے ذر یج کا کا انتقاددرست ہد :ا چا جۓے ۔( خناپیٹر اہ داي؟': ل ۶٣۷٣ء‏ بیروت ) ۱ 

مصنف نے اکا جواب دیا ہے :لفظوصیت استا لکر نے کے نیج سککیت داجب ہوجالی ہے لیکن ہوعت 
کرنے وانے کے مرنے کے یعدہوتی پان لے زماضہموجودہوٹش اس کے ذر بی ےقایت اب ت میس ہورتی و ا لف ۱ 
کےذر یئ فکاں کامضنہوم زمانہمو جویس م ایس لیا چاسکتا۔ 
ا توال خرف ےثہادت 0ا کایان ۱ 

حا ک وت میس اگ ری نے ای کش کوثورت کے ہا ںآ تے جات دیھااداوگول ہےگھی سا کہ بر ردگوررٹ 
آچی یش خاو وی یتو ھن سن دانےکو جا ہ ےک دوا یوارت کے ای مر دک یدگ ہون ےکی شہادت دےاگر چ 
ان ان کےا ناس ن دنکھی ہہ( خلاصۃ اتال کی ”بش ۵ کوٹ ) ۱ 

اک نے مردثوت کوک مکان مس رہ دیکھا اور نو لس یل میں یی ار لف پایا اس کے 
ان ددفول کے کا کی شہادت دی جات ہے ۔(ف وی قاضی خان ء ع ابس ۸۵ 1بکحق) 

گان رکرتے ہو ےکی کہم نے لوگوں سے منا ہے بلک ن اکر یو ھی ہد یک ہم نے نا ہو ےنیس و یکا 
لن ہارے اس یں پور ےک( دد ول میاں یدگ ہیں ) تام صودتوں می شہادت درست ہدیا تو لک 
ار رآد ہام دنیررو نے تر اردیاے۔(درفتار ٣‏ ل٣۹‏ ءرٰ) 


















می کلسوعآیائکیں 


7۶ و ٭ یا اود کیک عو جو می کیو کے 
2 خنن لا سر ود رن یں بَلْیْن ہت : 





2 کت تو‎ ٦ 


3 
٠ 


ا ا ا ا کا 
ہوں پا ایک مر دواد دوجس ہیں خراوودعاو گی ہوں ماعاولل ن ہو لان پرخدقرف چارٹی ہوٹگی ہو_ 


فماتے ہیں: مہ بات جان لو! میس سی سٹو یس : 


ہے :ضر فگواہو ںکی موجودگی می :ڈیا ہوسکنا ہے ۔ ی ردایت امام ما لن علیالرحم کے خلاف ججت ہےکہ وو موی سے 
جھاے اعلان' کش رطاق راز د نے ہیں ۔ائۂ بارے می ل1 زادہو ےکا اختبارکرنا ضروری ہوا کین فلا مکی شاو تک یکوگی حیشیت 
ٹین ہوتی کیوئکہ اے ولایٹ عاص لی ہوئی۔اس می اعفل اوزجلوخ تکا اعتیا پارکر تھی ضروری ہوا اکیونکہ ان زوفوں کے اخیر 
وا یت حاصل لیس ہوٹی سلرانوں کے کا میس اسلاممکا ابا رکرنائھی ض روربی ہے بجی 
یں د ےا 
شر ڈگواہوں تین کا ان - 

علا مہا نچمودالا بر تی فی علی ارح کھت یں راج کا اکیشر دای لے سک یک رہل نف مایاگکڑائی کے 
:فیا بیس ہے۔اوراگ۴ اس پراغت راخ کیا نیا ۓےکہرییعد بش شر واحد ہے ۔ تھا اف مان تھے تر 
السا معن ولک وَزینم“ے ام ےجس یں رواحد کے ذر یش صکرنا ا رئیش ہے۔ 

تھ الا سلامنے ا لکاجواب بیدیابے کر حد ینہ مشھپورے جرام تکوٹی ہے لبذ ا تساکواصت نےےقو کیا ہے .لی 7 
ہے۔ انی سک درست ہے۔( عنا شر الجدای ٣تل‏ 20 


ل۶ک 

















سممععسطا ٠‏ جا ھرمامعطان) 
اح می شر کرای وت مس اعارمشگایان -- ا ۱ ۱ 

ثیا کے وت ہنع رر سر کک کا یا ا شا نی بت 2 
زم دوگواہو ںکاہونا شضس رورکی ہت ایآ مد ہاگ رکوئی متا ز کٹا ہو دفو ںگوا وا اکرداراداک رکیل تج 

( ضرا ینا ے دای کیل یل را دیو کے 7 
بی یں متتا۔( واننلن یی 5ئ 2)۔: ِ 

(۴)حضرت عا کش شی اع نہ اوعاش دودیا خی وا روا 0 - 5ئ 7ا گیاہیں 
مس عزاا تگمیاشرط ہ ےکہ ذو ای ھکر دار کے حعائل او ہہتبین اخلائق سے متصف ہوں + ای طر مرربرست کے _ل بھی ضروری 
ےک ہوولڑ کی خی رخواہی کے جذ بات رک والا ہوججی اک نحخرت این عباس رشی این ما نے فر ماک دو عاد لگوأہاورخیرخواہ 
مر برست کےاخی رثا فیس ہوتا۔( مصنداماماجش250ح 1) ۱ 

)۳٣(‏ ضر تعمرریی او عنہ کے پا ایک معامل ہلا یا گیا یٹس مل مکاح کے وقت صرف ایک بمرداور ای فکوز تگواد ےت 
انہوں نے فز مایا خفہ فا ہے ہی اسے اتیل ق ارد ےتا اگزریش وہان شیک وت تو ئل رج مکی مزادتا۔ 

( حر طاامام ما نآن1:2535) ۱ 

(۴) ہعخرت ان غپال ےر ذایت ےک سول ال شی لہلم نےفر ‌کكک+كوھئئیئع)0۸( 
یا حکرکی ہین وسف بن مماد کے ہیں کی بدال نے بیع یٹ ای رکے باب م مرف اورکناب اطلاق میں متو لق لی" 
ہے.(جائع تر فری ڈگ الد یٹ ۷۰۶) 
شہادت نا م شفقماءکوذ ور بن کےاخلا فکایان . ۱ ۱ 

ام ری علیہ ارجم اپی سد کے ساتق کھت ہیں رعدالای اے سعید سے اور دوقادہ سے موقوفا رای تکرتے ہیں پھر * 
اک دک یا بھی روا تکرتے ہیں بی ےک ئن با لکاقول ہےکرانوں نے ف ریا گواہوں کے ایر 

ا کی راوی سی خرہ یر ےب ائی کش موق فاردای تےکر تے یں اس باب می ئمران صن مالس راورائ یرہ 
سےٹگی ددایت ہے نلاء سا ہہت تین اورومگرعلا کا کی پیل ےک اق رگواہوں کے کا ٹنیس ہوا سلف یں ےکس ی ان سنہ 
نی اختلافیجیں۔ 

: لا :متا خری نکی ایک ماع تکا ال میس اختاف ہے پھرفلا کا ال نل جس اتتلاف ہ ےکا رای ےگوہ دسر 7 
ُ مو سی کس کا نکاقول ےک اکر دوفو ںگواہ بیک وقت اح کے رقہوموزد یں 
8 اناج جا نیل گنس یلد یھ کھت ہی ںک ارد دوینوں پیک وت مو جو دنہ ہول اور کے ہو روگ ےگوایی دی تو میں نے 














فیوضات رضویه (جلثم) 
یش یکا کااعلا نکیاجاۓے مالک بن ال سکا بجی قول سے اوراساق بن ابرائی مک بھی بجی رات سض ای لم کےنذد یک 
ا لیک مرداوددڈودن ںکاگواج یککائی ہے .امام اہ اوداسحاق ابی بجی قول ہے ۔(جائمح رظ گك١١٠۷١)‏ 
ا کش ردولا یت کت لق اما تی 

جفرت عائکش سے ردایت ہےکہرسول ایی الف علیہ ول ہوم نے فربایاتم لوگ نیا شی رکروا سے سروں می ںکیاکرو 
او را کے وت دف بھا کرو ببعد بی ٹ کن نر جب ہے کی بن میون انصار یکوحد یٹ می ضح فکہا کیاکی ین میمون جھ 
ابن ابی نجیح ےی ردوای تکر ت ہیں ددالقہہیں۔(جائع نرک ۷ون ار یٹ ۱۰۸۹۰) ۰ 

جحخرت ابو وی سے روایت ےک رسول اوڈ ٥ی‏ ال علیہ لہ زلم نے فر مایا وی کے بغی انیس بوتا۔ اس پاپ مل 
تفزت عائش ای نع ہاب رابخا جمران صن ءاورالس شی انج امن ےی ردایت ہے۔ 

ید وموٹ 





شبادت لاب برا تما ءکااما ٌ 
رت ان عباس سے ردایت ج ےک یمکرماسلی ان علیہ زلم نے ف مایا کوٹ ز ناش تل 007 
ہیں کرت یں ا ددایت کے پادے مل ذیادہ بات بین کہ بیتفرت ای عبال پمولوف ےشن حضرت علیہ 
لمکا ارشائشش ہے پیخھدحضرت این عا کاقول ے(تزی) 
نیا کے ہونے کی حشرط می ہ ‏ ےکددوگواہوں کے سا عق ہو چنا ای حدیث ےلگ بجی خابت ہوتا ےکز ار 
مگواہوں کے پوائع یں ہوتا تا ان کابھی بجی مسلک ہاو دیھا ردان ےکی می منقول ہے۔ 


نا کی رانک اش نی بجٹکامیان ۱ 
علا ولا والد رض فی علیہ ال جم گے ہیں ۔فکا کی چنٹرا ئا ہیں ۔جوددر زی ؤں- 
(۱) مال ہو ۔بجنوں یا ابجھ بی نے یا کیا ضعقحی نہ ہوا۔(٢)‏ جاوغ۔ ا باغ اگ رھدالا. نے منعقدہو جا مۓےگانگر 
ولکی اجاذت بے وف رےگا۔(٣‏ اگوہ ہوا ۔ ششک اجیاب وقبول ددمردیا ایک مرداور روگورنڑل کےا سے ہہوں ۔گوا وگ زار 
. عالیء با وں اورسب نے ایگ سات ٹیا کے الفاغاضے ۔بچوں اود پانگو ںکیگوای سے ڑکا ئ یس وکنا فلا مک یگواہی سے 
اپ يامکاتب ہو ۱ 
مسلمان مردکا دک الما نکورت کےس ات ہےتگوا ہو ںکامسلران ہونا بھی رط ہے الف ائسلمان مزدوگور تکا اح 
کافرکی شبادت ےنیس بب ویکنا او راگ کنا بی سے ملمان مر دکا ا ہوق اس نیا ک ےگوہ ذتی کاخ ربھی ہو یھت ہیں کہ کور 
کے نہب کے تل گا ہو ں کا ہب +و :خلا کو رت فرانے ے او رگاءیورگیاگُل ۔لریںا اگکرکافر ماف رت تد ہوا ۔ لو یںاگر 














فیرضات رضریه ۷ث جتھ_... تشریحات مدايه 
اکا ا ماگ ا جات سے باپ نے ایک کے سا سے پا کرک وت مقر صوجوٹی ہوکیاوری نیس ۔ یو ہیں اگر 
عورت نے کواپتے پکاںکاوکی لکیہ نے ایکٹش کےساتے پڑھادیا اکر س یکلہ موجود سے ہوکیادرنننیں ۔خلاصہ مہ سے 
موک ل کر بوقت عقدمو جرد ےت چک رکیل مقکرر ا ےگ رسک حا رقرار ا ےگااور و کا کر یضردر ہ ےک مگوای دتتے 
وقت گر ولیکل ن کہا نے پڑھایا اذ شہادت :امتبولی ےک یخدا ےش لکی شہایت ہوئی موی نے اپ باندکا یاغلا کا 
یٹس کےسا سن اح کیا و1 7اد ک وا دوواایں سے کا ںکی اجازت دےدگ پر أ سک مو جودگی یں ایک 
شس کےسا سنے ہیا کیا ہو جات گا ۔ل(درمتار تاب الگا ءر ٣ل‏ ۸۵ء بردت ) 
نا ںگوا ہو ںک مو جودکی ہنفی راہب ارہیر . ۱ 

لس ا وو ای وت وی 
اوردد ماد لگواہہوں کے اخ نیا ح یں ہوا" 'اسے امام پابئی نے عمران اورعا کش نشی اتا یکنہماے رواج تگیا- 

علاماہمع ف امد رم اش دکتے ہیں ":دولما نگواہوں کے بقی نیا یس ہوتاء چا سے نماونداور جیوی ذونوںمسلرالن 
نہوںء یا کچ نماونداکیاا اسکمان بوامام امہ نے می ویا نکیا ہےءاورامام شا فک بھی ایک تقو ہے ۔کیوئکہزسو لک رم اش 
علی لم کافر مان ہے ": وک اوردوعاد لگواہوں کے ایریا نہیں ہوتا.(ایشی (بعء 7 بس 7 ءروت) 

جا ہم شبور ا بن رشدان کھت ہیں 

مامابولیف ام شانی ادرانام مالک ال بات پتفن ہیں بگواہو ںکی موخودگی اع کے لئے شرطے ےلین ان کے 
درمیان اس بارے مل اختلاف پایاجا ا ے کیا گا نال ہونے کے لئ ش مہ ےکیحبت کے وتت ا کی موج یکا 
عم دیاجا ےا ایا کات کے لئ شر سےکلقد(یشنی ایا :قول کے وقت ا سک مو جو دی کم دیاجاۓ- 

ان جنرات کے درمیان اتتلا ف کا بذیادی سیب ہہ ہے: کا گواہو ںکی مو جودگ یکوئی شری یم ہے؟ یا ا یکا 
مقصرباۃ ای الا فیا منیود خر کی طرف عق کےا ا رلاروگتاے؟ 

شی حفانن نے ار شر قراردیا ان ند اہو کی جو ما سک ہدنے کے لے شیا ے 
دش رات کیک ا گرا موسر فیا لاف سے پت پان نز دک یا گیل کے لے شر 
ہے۔ 

این رشھمدع بدککیتت ہیں :اٹ راورایک اعت کےند یک گواہ زا می ش میں ہیں" نححت کے لے اور نہد 
یکل کے ۱ 
ایا ےی لے ان ہوں ن ےگواہوں کے بی نا عکرلیاتھا او پچ را کا 


جج .۰ 











فیوضاتِ رضویه (ملتم) ‏ 
اعلا نکر دیاھا_ ٰ ۱ 
کر ٹہ 7 لے 
ام مان کک ول بی ری کا ان ہے اس اع کااعلانکرواواس یس (اعلان کور )دک بیز 
مصف نے سابقہسطور ج لکواہوں کے لے جوشرائ یا نکی میں اب بیہاں ان کے سج بک دضاج کر رے 
ا یں سگواہو کا آ زادہون اس یضر وری ے ے یوک فلا مکوولا یت سی دومر۔ رے پوکوئی زا ذکرنکاافقیازکیش ہونا۔ ای 
ط رح تقل من دہون بھی ضزوری ے کیونکیگوئی ال یادلوانی دوس زے پر کیا اپ اونگ یکر ری طو بے نافذنہی کر 
سن ای رع باغ ہنا بھی شر ےسیک :لغ کی دلاین شر طس تی نول جیناکرمعنف نے خودا باتک 
دضاح تک ہے ان دوفوں لعف اور یوقت کے شی ولا یں پائی جا مگواہو ںکامسلنان ہنا ان لے شرط سے 
یی ای صدن* 7 پا گذائی یس در ےسک اس پھ نے لوط“ ض کا ھطئر پ ایا لکامفبوم یہ ہے کو یکاق زی 
سد مور تھا و ات 
مگواہو کے رئا عدم دص فکابیان 
لَيْتْمَرَط وَضْف الدكُرْ وکریٹیاینشز زرَجْلِ وَامْرَاتین 'وَفيْي اث 
می رن الال , رَمَعَكِِْث فی الشَّقَاقاتِ ِن قَءَ دای وَلَتَشْتَرط 
الَْدَالَةٌ تی يَتعَقد بعضرَۃ لاق نک جَطللتَاليي رَجئۂ الله .لہ اق الشَقَءَة 
.ماب الْكََامَةوَاْمَاييق ِنْ اَل الِمَاَق لم اه نال الا فيْكزنْ نآ اي 
المَهَائةِ ٤‏ 
وَهٰذا ال لگ عم ازع تناید لا زم علی کر لین جنےبہ 
لع فِ بن آفل ِا 











را مع لد َسْلعتْيَ رك میڈ ۔وَالْمَحْدوذفی الَُ 
کون آفلِ الدّهَاموْتَعَ: لوٹ وو هي رہف بی 
زی گنی ماد سيا بی العقتني . 

٠ جم‎ 


) مگاہوں کے لے)ذکرہونےک شیا از کگا سیا یت ککہایک مرداوردوگورنو لکی مو جو ىًّ بھی وا 
منمقد وکنا ۔اسس بارے می امام شال کی را علف سے تتقریب تشبادات کے جاب می او 7آپ 


سے 











فیوضات رضویه (جلاٹم) 





بے ات ان لی گے ہی کے لیے عدال تکوش ۳ قرازیں گیا سڈ وو ٌ 
زین با ور یک جوا شا یکی زا ےک فف ہے۔ا نکی دییل بے ش مز تالق اعز از کےساتھ ےاور اک 
2 ات کے لاکن ہے .نجار دن یر :دودلا یت کا رکتا ےت ووشباد کات بھی رک ہوگادہ ال طر کہ جب دہ 
اپےاسلا گا ےک ات پتھرف ہم دس یا دوسی دوسرے تصرف ےگ رد ری بڑا کیونکہ دی 
(اان کے اتا ےا ددصر ےکی ما کے نیز وکرین یی لات کت ایب ملایح 
بھی رگاس یر ورای من کے 

جھ ئن پیعدتف جارل 97 شاودرتا کات بئی رکا ہگا۔اس سے ادای 
شبادتکاش وت ہو جا ےگا 'اکی کےا جرکی و سے ہو خوالیمافعت کے باخ ضا اس بات سفت ہد نے :ای کی 
جا گی جیا اکا یی پافرقن کے بیو ںک کرای مایا 
نیا ںکیاگواہی بر وص فت کرش اہب ارب . 

ےت سے و و نو ا مت 
شرط ہے لہاان کےاذ دی کعورت لک یگواج یھی الاطلاقی درس ت نیل ہے ۔ بجی احاف کے نیک ا ہو سے گا 
گی یا یش تائ قول ہے۔( اہب ارہ ٣‏ ۳۴۹ ءاوقاف باب ) ۱ 

اع مضحقد ہون ےک حرط مہ ہب ےکددمردیا ایگ مرداوردوورٛیں عائل با اور7: 0-0 ۔(د نار تاب 
لشکاج یر راک میس ہے فلا نعقد بحضرۃ البید والصیانِ لا مو او زیو کی موجو: رز ےلاب‌ہمنا۔ 

رہف 
فی نکاجکس ڈیا شی شاہ بن کے سا نے ون ےکابیان 

علا مر این شا تی تی علیہ ال رح کھت ہیں زم ہوا ہوں کے زی وکا متز ہنا ردری سے تا اشک 
جات ولاڈلمی شر ہے لیا اراس میں نقاب بجی نکر حاض ہوق فا می ان سکی رف اشمار ہکاٹی ےا اکچ چر ھا رب میس 
اہ ہے اک راس وانے ا یئور تک خی تکو ہد پا یں او کھرے بیل سے ا لک یآ انار ہے ہوں اکر ٗکرے مل 
یی ہو ا با ےاداگرای کے اتکرے یئور تی او کی شی بای سے ۔اورگرد ود تر 
میں موجوڈیس اور نکی آ1 وا زنگھی میں چامحتی ا سک رف سے ا کا ماج ول۸ ہوا ابر 
اح ی کو تکاام ذکرکرد نا انی سے جییگواہو ںولم ہوک وکی لک مرادوج یکرت ہے- 

اک رگا وا کو ہی نے ہو عورت اس کے دالداددا دا کنا شک ادا ماف ے٠‏ کر 

















فیوضات رضویه (لمث) 
بھی جائ کا سے مطلا ایک عورت نے وکا حکرنے ون ےکوگواہوں کےسامئے اپتا اویل بنایا ہوقال سے نکا حر والالو کے 
د ےکی نے ا نعمگواہو لکی مو جودگی می اتی م کلک کا اپنے سات کرد بایایو ںکرد ےکم ن٘ کورت نے مشھے ان لیا کا 
: تار دای نے ا کا یا اپ سا کرد طر بھی دام خصاف سو برا وا لا شی خاں نےفریا 
کرخصا فکا عم بدا مقام ہے ا کی بات پنل جات ے۔ اور کم شید نےپھنیہعھی یں خصاف یق لکیاہے اور 
نادیم پفمرات کے جوانے سے ہےکہ پہلاقو لچ ہے ادراسی برفٹی ہے_ ب می فضوی اور وی لکیپصل یں یی اک 
فو بش قاقرار دا وک خصاف سکقول لاف ےا اکر چخصافکابڑائیمقام ے۔ 
(رواج رکتاب الیکا رج ٣‏ ب ص۲ ۲ء داراحیاءالت امت اح یردت ) 


شارت نیا ش اتی ای لکابیان 

عطامدائن دنا می خی ال حم کھت ہیں۔ 

الاسلا تا رزادد ۓکہا ہےکہ اس وقت چائز ہوگا جب دداپے ئل ہوئے ھی رکرےمن لن نے لا ریا ' 
سے میک ناکرا نے ناب ہوئ ےکا رکیااود فیا حکردیا ھا بیکا ٹین ء لی اگراس نے ''فلاںعورت سے نیا ںکرلیا ١‏ 
کہا ہق وہکاٹی ہے اوراگر یو ںکہاکہ ٹس نے فلا عودر تک اپنے سات نا ںکردیا نذ کال نہ وگ کیونکہ اس کین یس دوناب 
ہے۔ اود ہرایرگی دوعپارت جوائجگی ؟ جم نے کرکی ہ و وا با فی مرج ہا ونس میں بھی ا کرای ترجا ا 
ال ولیۃ دای فی کےحوالے کی ہے ۔(ئ الف نالوال النکاع رت ) 
مرا داجہارگی ٹا کے انعقادیں مرا ہپ ار نع 

علا مم عبدالرتن جز ری یھت ہی ںکراترار ہکا اس مسنلہ می انفاقی ہ ےک دکے :اتی کےطور رئیا مق ہد اتا ہے۔اپڑا ٠‏ 
کوکش کسی سے کک ریش ان یٹ یکاعقدقہارےساتم کرد یاادرددتقاعطب ک ےکم قو لکرلان یا ہو ےگا ۔اگرچہ 
دوفو نے ہہ بات نراتی کےطودر بی ہوادرطلاقی دای میں یی ہے۔ 

جا زززقکریا جچاے اس متلریائ لا کا اق ہے دوفریاتے ہی ںکسیٹ کوو رکیاجائے اورال رح دب2 
ڈالا جا ۓ مج ںکوشرگی طود پر جج ر(ز برق کچتے ہی سکیس نے فلا ں کور تکا مکاح اپنے ساقحقبو لکیا ےق زتاح منعق نہ ہوگا 
اف اس سے اخطا فکرتے ہیں ددف مات ہی سک ججری طور برا کر وا لی عق ضق ہو جا ےگا 

( تاب لفقہ ء۳ :ل۲٣‏ ءاوقاف ماب ) 

ولا بیت کا میں کور تکیححقیت . 
حخرت ابو ہر کے کی ا لم نےفر اکور تیاور ت۷ا اح کرے اور تگورت شو اچافا 


کپ یم 




















فیوضات رضویه (ییٹم) 
کر ےرود ددرت ذ نال بنا ربتی ہے جوا نا ناج خووکرقی سے( ان ایرمنگو و شرویف: جلرسوم:عد یشنم ۳۵۳) 
عور تی گار تکا نار نکر ےہ کےئز و یک ا ماد اتل اق عورت سے ےج سکو وا یت عائل ش بد یا 
پھر یی تی گول ےکی اچ بالشکدبیانقیارحام٥ل‏ کہ واپنا نیا اہ ول کی اجازت کے ٹف خو کر نے یا کی 
انا کیل جنانے اس یا ما وکردرے چنا نیا ری عورت کاو 
موجود ہو ال گور تکا ار یوک ناب ہاور بات پھلے ای ابی ےرس ےکوی بھی دی موجودتہ ہو رکال 
شی ہوناے۔ " : 
ہذاحدی کا حائمل یہہ اک ہپپتراورمناسب بات ہہ ےک جم عور کاو موجودہوق کوئی دو ری عورت ا لک ناب نہ 
کمرے ہمد وو یو کر ےاوراگمر وی مو جودت ہو کل رقاص یکو ولایت حاصل ہوگا جوا ل کور تکا نیا حکر ےگا ۱ 
ارت خودانا ا کرے فی ہ کے نزد یک مرادیہ ہےککوئیعورت اہن وی کے ایام نہکرے ۔ ال طرح عدیٹ 
کے خریی چملہکا مطلب نکی مدکی شی مہ ہوک جوورت ا شوہ رسے مومع تک گی ٘س سےا نے ای رگواہوں 
کےاورال کے یکو ہو نے کے پاو ہو دتیاح کیا ےتا کی عمامعت زنک ےعم یس ہو اورحضرت امام شا فی کی مرادکی ری مل 
بیمطلب ہوگاکہجوکورت اپنے وی کے بی رابنا کا ںکر دہج ب بھی اپ ال شو ہر سے میا مع تک پگ یگوباز نا کاارنککا بک بی 
انام شانلی کے نز دیک نس طر کسی مور تک ا دوسرکی عور تکا عق رکرن ےکی ولایت حاص نی ہوتی ای طر حکوئی 
عور تخوداپنا عق کا حر نے کاچھی اخقی یں گی چنا ٹوا کے ہا مور کی عہارت کے اض نا ہیں ہوتا۔ 
مارثہاد تکا ییان 
. اگ ج دای کیچ خارشن نے نمی اریپ کا ایک ف انان لکیا ےجس سے رفابت ہت سے گواہو نکی 
عزتافزا کی حا چایۓ- 


احطا اویل رے: 000 "0 ا 


کرکتاہےاپنامی ظلام ڑکا یا ںکرو سا ہے جب ددولای تکاائل ہڑگاق ا ے شہادت ( کرای ) کاھی ائل ہونا 


چاتا۔ 
ال ایک سوال ہے:اوردہ یکا رن کل و ولا یتگل ہو جا ۓ 
لاد نکی شہادت ادراداے شپادت ددق کا تقرار ہونا جا ہے ۔ اک کے جواب شی معنف نے یہ بات وا کی ہے: 
نخس اوقات ایا ہکن ے کگی شع شہاد کال ہز ین اواے شہاد تگال دا 
ا کی مال ىر ے :ا گرا کےگواہوں میں ا ہیف موجودوڈافرقن یی ے سی ای کک امو جدہ وم بی 








فیوضات رضویه (+ٹ) ۸ ۸ 
ہے: فیاح مضعق ہو جات ےگا ک کہا ینان اورفریقین میں ےس یکابڑا شہادت کے ام میں ین اکران دووں کو ٭ 
عداات می شی لکردیاجاے نذا نک یگوابی ممتریس ہہوگی یوک ادا شہبادت کے اب یل ہیں 
یکم عدقد فک مزا افش کا ہے یکا کے مکی و نےشری ممانعت کے باعٹ شہاد تک ادا )ا 
شمرفوت ہوگیا ہے لین ا لکیف وگ کی پرداویی کی جا ےگ کی شی انت ام خادت کے ساتویں ہاور 
1 اپ اص کےابارے ون تی شہادر تال شار ہلا ایل اس کی گوای مر کا درست ہوگا۔ " 
ا کے اتا ضردرتذزبان کے تو طکایان ۱ 
علامہاہکع قد اصدرجم او کک ہیں " :جع پان ض جات ولا ۷ا ھ7 کیوکہوداور 
کلذ انیس جا تاس ب ےگ گےک یر ددساط ہد چا شگیءاے ا کی ضردرت ہ ےکردوا کا ام لعل ے, 
اس طرح عیشت ہو جو اتا کے لیےائ سے لا ری مھت وی 
نہیں۔ ۱ 
اس یےاگران بیں سے ای تن لج ول ا خاوندٹش ےکوی یکم رب اتا ہوددھ لی می الفاط کی اورجیں ' 
ا تادداپ اش ءاداگر دفو ہی ایک در ےک انی چان وا بات کش درت ہکا عم ہوک 
دو رڈ خی ک فادہا ہش ا ےکوی درا عائٹس جائے جودڈول زا یں جات ہو ۱ 
(مٹی کاب الناح) 








00 

قَال.×لاَانْ تَرَرَج مُْلِم ذِوَة ذيعَهَاوذ تن جار عِنَة ابی عَییْقةً ٤‏ اي يُوْمْف .وقال ۔ 

مُحَتَڈ وَزْقَر ا رز .4ن اسمَاع فی الیُکاج حَهَاكةوَلَمَهََةَلِلگافر لی 

الْنْل َكانهُتَا ما لم يَسْمَعَا کلم الْننْظم . 
وَلَهُمَ اَم الكََّكَةً ة٤َشْرگٹ‏ فی گاج عَلی اغیبار ال ات ال لورُرهو عَلی مَعَلِ 

ذی حطر لا علی اتا جب المَھْرإِذلا هَهَاكََنْنْتَرَ رط ِٰ لُژوم الْمَاٍِوَمُتا 

شاصتان عَلَيْھَا ؛ پحخلاف ما لالم يَسمَا کلام ازج لن الَفة يد کلامم 


وَالمُهَادَه ضط عَلَی الْعفدِ 











َ< رے_۔ے۔۔ 




















فضات ×ط و 
فیں ات رضویه (بلام) 


جم 


ری سان روزیزں اک کو کے رای زی عورے کے سا شاد کر لے ق مم نلم الوضی امام 
اولیسف ک ند بک بدرست وکا ما را 


ا 

. اما ذف ریف مات ہیں :یپا ئزنڈیل ہے کیوکہ( نام اییاب دق لکو)ضنادی ْ : 
گرا جاان را لا لااو د ےکا کان ون نے سلان ام حائوای مان ×ش 
رات( تن کی ول ہے :لا می کیا یڈ راس لی رکھاگ یا اک 'اخات لک کااقبارکیا جا گ ےکیونگ :ایک 
ہار دک اجتلا ام ہے کی راہ رکے دجو بکا انار کیا جات کیکنہ مال کے لازم کے جانے کے بارے 
می گوا یکوش یق اناد اگ ذو دفو کاو کورت برا وہوں ے 


کرد صسودتہی کے لاف م اجب ان دوول نے شر کلام تی نما یکر زان وڈ فریتن کےکلام 
: کےزر بے تقد وکا ورای تر پر 7 لے : ۶ 
شا سل رک شہادت میس اسلام کےیشرط ہو ےکابیان ۱ 
لا عل لی نمی عل ار کھت ؤں سلمانم دکا یا مان گورت کے ات 7 گوانہوںکامسلران ہوا ایر 
ۓے :الما مردورت کا نا کافرکی شہادت یں ہاو رکا ےمسلمان م رد ماع ہداس نیا کےگواو زی 
کافرجی ہو یں اکر چکارت کے نہب کےخلا ہما ہو ںکا رپ ہوہلا ود ت خشراضی ے ارگوا یہو ہپنگں۔ 
و یں اکرکافر وکاف رکا گا رؤا کےکوا کاف اہ کت ہیں اگر پچ ددم نے خمہب کے ہو ۔جودار یچ یا فلام کے 
مان ا ہوا ادس ا دول وی تھ ج ٹا ےکا بسک یں پزوہ بہ ان کر فلامآ اہو کے پعراںل 
نیا ئک واقیادی کہ مارےہا نے کا ہوااورال وقت ہار ےسزا اٹ اودلو بھی موجودتے بش نک یگواہی سے کیا ہوا 
قؤنکیاگوائیٰ ما نکی جا گی مسلمانکا اذہ سے وااو رگن تے؛ اب الما نے ما سےانکارکردیا تا نکی 
گواچیٰ ہے نیا بت تہ ہوگاں۔ (درمتا تاب للاع) 
ایجاب وقو لگواہوں کےروبروہونا ٠‏ : ' 
نظام الدب تق افتہاراحاف ےق لکرتے ہے ھت ہی کہ بای توق دافقیارا کوکخوط رک ےکک ارک در 
گیا ہو ددردوں ایک مردد ود کاایباب ول کے دقت بدا شرماناع ہے لوا ہو کا عائی ان ہی دی سے و 
ودای ضرودئی ہ جےگرسب نے ایک سات نا کے الفاظ نے اورمساران مردکا فا ہمسلرلن قورت کے رات ہو گواہو ںا 
ملمان ہو بی شر ہے۔اپذرامسلمان ردوعور تکا کا کافرو ں کی شہاوت ےئیل ہما ہاں اگ کاب خلا نھرایرے 
ملمائغ مردکا نیا ہوا اس شیا ک ےگواوذک یکافریھی ہو کھت ہیں 











[یرضات رضریه(طم) 
کس رہ کے 
ووالفاظز پان سے اداگر سے ہیں اگ نان ک ےئوس بت فا ہدیا( نیرک تاب الگا ) 


شیا ت شا می زی نتم 
ال پیل ہ بات دا ہو ای چا ہے یا ا و 


زی ہونے کے لی بات شر یش ہ ےک ا کاب می ہوبگ یراق لکیا یھی شکیرۂاورگویچھیاڈی بن 
یت ہیں لیکن لا نکا نا ڈو انرک لود ت کے سای سناس عبات شذم ارت ےمرادائل 
کتابفارتہوگی۔ 

اامحراوراام زفرنے انم فک تاذ بی دحل مین کی ے: :نا نی اہ یکا مطلب ف رن کے کمن 
ہےاوکو یکا فی ملا ن تفلا گرا نہیں در ےک "جاک ساب سورس مصنف نے ا با تک وضا کی نے 
مگواہوںکامسلمان ہون ضروری ہے۔ 

اما مجھفرماتے میں :اس لیے اگ سی ملا نکی شیا ذیکورت کے ساتحد نیا حکرنے کے دودرا نںگواوڈ گی ون اورو 
دوس فرش نکاکا مک نبھی لی قگویاانہوں نے مرا نکا کلام نائینئیش اس لے یکا منخق زی ہوگا۔ 

امامابونیفراوزامامابولیس فکی دیل ہی ہے : لگا طسوا یکوش ال ےق رارد گیا تاک لیس کاب تکیا جا 
کے جو ایک ایل اترام چز سےےجلقی ہے کون یف رداج بک نے کے لےمشرد ذو کی ے یکا لازمکرنے 
می شگوای ش می گی اس لیے بیگوامی کور ت پرلازم ہو نے کے انار سے ہوگی بن اذا فور تکاگواوی نک 
ہے ہا درست ہوا یردب لام ہونے دای چک اداشگی ہے اورائ کاو جو بگوای کے بی رھینکن ہے اس 

لان دوفوں ذمیو ںکیگوائی'مسلمان مد کے خلا ف نٹ ہلوگ ایا امھ نے ج مکہاہے :رای ط رع ہوگا یی ان دونول 

گواہول نے شوہ رکا کلام ستا یں 

مصنف ف مات ہیں :جب دوفو ںگوا وش ہرکا کلام من بی نی ہیں ا سک یف ×تا چا جے:خقد 
فریین کےکلام کے ذر ہی تقد ہوا ہے اورائ سواہ یکوعقد کے لئ شمرطقراردیاگیاہے۔ 
شہادت نا شس جب عا لک بن انگاکردیی. 

علامہطل کال بن فی علا رح کھت ہی ںکا اک رفا کےگوا و لسن ہوں یااند ھھ یا ان تس کی حدلکا یی وڈان 
کیکواہی سے اح منعقہو چا ےگا گر اق جن میں ے اگ رکوگی انارک ٹیھےے ا نکی شبادت سے نکاح خابت نہ ہوگا۔ 


عورت ارد یادفوں کے او ہد ثحاح ہوجاے گاگرمیال پ پش سے اگ نے نا سے الا رکردیا زان 
' ےھ 

















[ فیرضات رضویه (طلتم) 
لڑکو ںکیگوائی اپنے پاپ یاماں ک ےت یس مفیڈیں,رمشلا مرد کے ےگواہ تھ او‌ثورت الا سے انارک ری ےہ اب 
شوہرنے اپنے بیو لکوکواہی کے لے بی کیا ا نک یگوائی اپنے پاپ کے لیس افی جا ۓےگی ادراگر دو دوفو ںگواہ 
وووں کے بے ہوں یاایگ ای ککاء دوس ادوسر ےکا وا نکیاگوابیکسی کے نیس مافی جا گی- 
(ددٹتا تاب ااع) 
سب شاو یل کے بارے م نی احام 
قال فوَمَٰ امَر رَجَا با برع کہ 
ؤاد یِوَامُمَا جار الیگامُ)4 1ن ات کل ات رَا لَْعتهِلابکادِ تذل َیَکُونْ 


سن رت اون ە 









یچ فر مایا جبکوئ یح کی دوس ےش کو مہ پدای کر ےکمد ہا کین ج کی شاد کرد ےا ورگ ونس ای کور کی 
شمادیککردے دہ باپ وہال مو جود+واور ایک وا کی موجودگی میں شادیکرے ججوان دوقوں (ش]شفی کی کے باپ اودر ا کی 
اد یکر نے دانے )کے علاد دہ وتو متا درست ہوگا- ۱ 

ا ںکی وج ہہ ہے :اس کے اتھادکی وجرسے با پکو بات خود عق رکردانے والا تا دیا جا ۓےگا ال عصورت مل (با پک 
طرف_ مقر کیا ہوا کیل سی ہوگاا یکر نے بوالا (یا یغامد یۓ والا) ہوگا ساس اختباد سے شاو یکر وانے وا گواوشار 


' وا لیکن گر باب موجو نہ وق ایاکرنا جائ نیس + اونگ خقلف بت الس رت می با پکو بز ات خود رک ردان والا_ 


نین رای جا تا 7 
ای بمیادیہ جب اپ اتی با مکی شا دا ای کگواوکی مو جوددگی می کر ےن اکر دو رکی سوجودم تو یئز گا او راگ رموچور 
نہ وو جا یں ہوگا۔ 


موک لی مو جودگی ہش ول کےا کا شر 


علام علا الد تی علیہال ریت ہیں 27 ےی ےیلےک افو ےکردے - 


























اس ےا ود ےت کا موجودتھا نو زاب ہوگیاٴ پاکہوودڈو ںگواہ ہد جال 27 
پاپ عاققراورموجود تھا ہوا نی اکر بالدکا ا ا کا اجازت سے اپ نے اٹ کے سا نے پڑھایداگر 
لڑکی وت عقد جوٹی ہوکیاورینش نی اک رعورت ن ےس یکواۓ لا ا کادگ لیا :نے ایکیٹش کے سا سے 
پڑھادیا لو گر موکلضوجود سے ہوگاورننکیل ۔ خلاصہ یہ ےکر ئل گر موق عقہ جودہ ےا اگزچہ کیل عقدکر پا ىیگر 

۱ موی عاق دقرار پا گااو روک لگوا ا بیرود ےک ہگوادی دی وت اگ روکیل ت ےکا دی نے پڑھاا از شہادت: 
ختبول ہےکہییقداپنیٹ لک شہاونت ہوک ۔(درمقار کتاب اناج 
گوانہو ںکا یکس می ہونے انی اعظبار 
تچ ظا مال ری تما احاف کش لکرت جندئے لت ہیں بک ای کگھرم نا ہاور یہا کوکش ہدس رے مکان 
می پھلنگ ہیں ج نکداخھوں نت ےگواڈئیس بنا پر دودہاں سجن ر سے ہیں ہاگرد ولیک انی دی ر ہے ہوں ق ا نک گوای 
متبول ہے ورننئی ۔گواہو کا یجاب وقول کے وقت ہون شر ہے فان 1باج اجازت پر موقوف ے اوراییاب وقول 

مگواہوں کے ساتے ہو اوراچازت کے وقت نہ تھے ہوگیا اور ا این ہوا تس مت یٹ 

مقررک لیے جاتے ہیں:جگسد ھا م حاض بنا یں جنضوں نے ایجاب ببول من اگل شارت ہیں۔ ۱ 


"۳" 
نون کےذر ہی للا حکرن ےکا گا : 


مف یح یبدا نقیوم ہار یت .ین کےذر یا کر ن ےکا کیب صپ 3ی ٛے۔ ۱ 

سب سے پیل پاکستان سے میا فا رم لی اورا نکال ف لکرمیں۔ جوف رلک سے باہرہے ٠ا‏ انام" پیداور 
اکر ےکی کافذات اس کے پا یں کاردا ارک ادا کک کے وہک ےکر 
ان جیوں کے۲ ۷ا نے اہ ران ک یصو کہ بر کرت ےکیلے عپاروں کا فار با سج ی۔وداے قُ لکر کے 
وائیل' دی ے۔ لہا کر یل کے اوران تو ںکولڑک کی تا ی00 
ریں۔ 

کی ییاں ےء اکا نام پناس کے وک لکا نام پا وی ہیانے کے دوگواہویں کے امو می اوران سب 

کے تظاکر و یں بچھرشا دی کے دوگوادہنالی :ان کے ناسحہ پت اور کرو ائیی ے٠‏ ا 

جب اجھ رآ یھ کے دوفو ں خر چو کا تسم ہو نے یی فون سیٹ کا خوان کے سا تن رس تام 
خلا ن کے نام فارم برک ج ہیں۔ اھ رے؟ ھی اور ھ سک بھی میک کہ یہ ایی ادھھرکے بیہاں اوھ ر کے 

.تپ لے 











فیرضات رضریه (ہِث) 


وا ساب کا خوان فارم اھر نے تد تی سے لیے والد 


کانام لود ینگ مل کر ےککھاا ں۷٣‏ أ ا ہد اے؟ کی سے ہےااود نوک کے ے؟ لی ےب" 


کنا کا دشار اہو فکا خواں ہاگ اک ےھ 12 نا ہونے جاہچتا یت اک ددم رن او کو ین نین 
بٹکا ہق ہا لکرنےاورناح پا گیا دےد ای ےا ے“ ےگ کا یا کی ون ے۔ 

7 کاو کون ہے وہر ںا الک سے اپاز تن ےکراکیلرگیکا اڈ ےا بی ۔یاغون کڑس 

کا ہو کے مائنےایواب دو لکر ایی ای کے او تو سپ و گی 

فا کایکیاب دفو لکردیاجائۓ شون ےکارکل کرش نے فو لک تق مر ک۷ وس نات الا ےنت 

ان واہوں کےدہ رواپ فلاں مکل کےا کیو لکی۔ گی ۔ رون بر ہوا بندویست ہو فم ٹین ایک دو ےک 

انی اہو جاےگ سای ارہ تن پہومایاں ہو 


کون نے چا ول بجی وا ےا دا فا مل رای اکا یلاہ ودای ےد تنا مو جو دی جن ۰ 


کےدوواواوران ک ےڑج شی موجود یں اکا :اتاج ہوا 
۱ فان جب ا فارسوں کے مطالق ناما یتہ پاوددہ منف ری ےا نامک ہونے الا کے 





۰ پارے مل اجازت ددرضا مز ٹری رک اق رک تائید و ش٥‏ خی را ضا مو جودے اد دوس رکی طررف سے پپدک ا قیا کے 


ماقم ئل ٹکرالے ےو راہ لک موجودی ریا ڑکیا درستد ہل 

پر کون یفاکان ڑ ایوگ م کوک نے خ ام 
آے دن اریپ ے یں .کاب خوا نکیا مل مک ہیک ہکا ےاو یا نکی ہی شا دی ے دی ویش 
اتارک اف پک اددیرہ کک جب ا اک کا ش ظا ایا ہناے۔ 
لی ور ہے ہا کک شی ضف سے مکاح سڈ پآ ون کا ارک دی لی تد 





رت دحیات ہت سے ددم رے ام رگ ا جا پا ٹک ٠‏ 
ےکی شڈ مر سادا مو ا مرو یب ایا ا جودددمرے معاطات ٹل 
ان وی رد ے انتا وکرتے ہی اد شا ملا“ وہ یش رما جاک 


ے۔ 
نوع چو وو ٠٠‏ .: 
٠‏ فظر مآ کر لا پڑھا انا ا جم ور 0099 ورای 
















فیوضات رضویه (+كٌ) : 
سای سےفرا ڈکیا جاسکتا ہے۔ضلا نکا خوا نکولڑکی ا ےا رید کا لاک رش 
ایلوا جال ہیں ۔اگر لی خان چا ہیں کس ڈراو سکرس ہل سی ہے؟ ما خوانئیس جا تاس نے _| 
لا رثا کااجازت دگی ہے پان پائٹ پراسے ا لکیپھینخی س۹ رک ر کن لوگیں کے علادوکوک یل جات اح 
پڑ ین ان ےگوپچگھلوم میس ۔ دو ہریات شی اب خانہپرا وک کےقم اٹھا ا ہے۔ یہا ںچھیلکن ہشن کی نورلڑکی ٠‏ 
کی دکھائی اور جیاہکرکوئی دوسری دیدگی۔ مکائغ خوان ان حقالن سے ہے ہے۔ براددایا دونرکی اق لگا ھن دالا 
یں جا تا یگل ائل ان پرانقیارداختادکرتا ہے اور ا سک جیدر بھی ہے۔ بای ہہ ہرددڈ تقر یپا وگ شکوئی اح 
آ تد تا ہاوفا خوا نل١‏ اٹل انہپ را اوک کے جچملکوائ فک مرک رتا ہے اورنکا پڑھاجاے نلیا وفراکاریان 
بھی ہوتا ہے .تا ہم جہا تک انسان کےا اہ ای لاگ ہے۔ اق سردخدا۔ ون نی مرکودہ الاظ رق پاظار 
کےساتھفارم نل نے جانمیں فرلقن می سے جوحاضر ہے ا کوئس کے والد من اور ونجراعزاء کے سا تال تق ریب 
یس مگوکرریی۔ 

لٹ یجن نکانا بھی ہشیت سے کا فارم لھا ہواہے :ان میس سے ولگ جوا کک اور شھرٹش رج 
ینک ای حاض ری اب ڈیا خوا سے ردان تک تاقرلوو کارا کر دا میں ۔ یصاخ ب ثافارم. 

. باتھ یس پک اورو اس رس جو فرب لکاالگ ہی ہے ا کا نا ولد یت پت ای سے دیاش تک بی ۔دد ات جا ۓگ 
آ پ فا پہ چیککرتے جائئیں ۔بچھردہاس کے دوسرے ایگ جن کے ملا فارم پ ‏ جخط یں ان سب سے ا ن کا نام پت 

ددہافف تک یی اورفام چچی ککر تے جامیں۔ دیکرشرائ یھی ان سے یں کے اورک سے جڑگیا ا ہرہے اکا نام 
معلو مکریں اور ثیاح ےمتلق معلومات اس سے پوچٹیں ۔ اس رح خام متعلقہ امو رکی دانع محلومات عاصل ہو 
جا گی۔ ہل ىہ بات گج ذ جن رہ ےکنا خوان دوط رح سے اییاب بقو لکرے: 

(ا) جہاں نیا خوان مجود سے وہاں لڑکا سے مالڑی اس سے اجازت اورشرائط نرہ با مشافہ ٹ ےکرے اور 
دوس رےف ربق سے بذر دیشحایغون بر مار ےکرے۔ ہرا ںآ دٹی سےٹایقون پدالب کر ے جم لکافارم کے او پر نام درخ 
ہےاور ا کی قائوٹی فی تک أس فارم پر وضاحتکرے۔ اب ا لعل مل ایک فی اصای موجود ےہ +دوسرے 
فرلقی سیون پررا لہ ہے۔لیوں اییاب وقب ول1 سائی سےکریکتا ہے۔ 

(۲) ناپ ھن کا دوس اط یھی استدا لکرے اس طر حکہجوفرقی حاضر ہے وونذ اصالے اییاب وقجو لکرے 
ایر جوف ری بیرون ملک ہے ءا سکادد کیل سکانام ا فارم یرکھھاہے+دہ یہاں سوجود ہے۔ لاح خوان ا نگواہوں 
کےزدبردشنکا نا مور کیل ےق رر کےگواان فارم پر موجدد ہے اس کیل سے نوں سی فلا ںڑکالڑکی ولرفلاں 








[ فیوضات رضوید (جلٹم) 





نت فلا کا ا ات تق مل مو ویک یا عندالطلب کے بد لے ان ران خعگواہوں کے روڈ ہت 
ےنا کیل یل ان شر کے ساتوقول ہہ دہ کک ہا قولی ہے جن بار( )اواب وقد لکیاجاۓ ىہ 
ایام ش رم ہو جال ۓےگا۔ پالفرن انی اعضیاطوں کے باوج دکوئی 1بہام پا لی ہوئی تو ا کا ازالہکیا جاسکتا ہے۔ خلا اتا 
تم کے باج دراو تو جا ے انپا ارک ایب :وی مز جو ےکی اور ےکردایا 


جن کوک بات تی ۔ دا وکرا سر ٹون یں تر ا ری ورپ ہمقرددوکیل اورکا ان موجوزد ہیں ان کے دکاتا کا 


کرنے سے کا ہوگیا۔ 


ار اکپ ےت ہدقہدے ہپ فا کا ریکل رب“ س2 
الیکا ازالن ے۔ 


۱ ٹاہ رکز بک بیافون مرکا ں کا 2 


میا ںکیل مز چا چیزد لکاہوناضروری ہے ہگور تک رضا مندی :ہس تک اجازت ہق ہبخْن اورگواہوں 
گیا مو جودگی ہاگ کور ارکان ددا جات اوشرا ناخ کے موقر سو جودوں و ناک ہےاصورت دن ریا درس تٹئںش 
ہوگا ون یا انرنییٹ ہپ ما کی صورت می گرلکی دانےاس با تک شہادت دی کہ دای وی1 ےجس سے اپ 
کا نیا حکرنا ات مین کا خواں ز رشن ایاب وق لوا ہو کی موجودگی ی کراد تاذ ا یمک لاح درست 

ہے۔صرف !تق ہوتا ےک ردواہا میاں خود مو جو نیس ہوت نین ا لک یآ وا زس جائی ےہ سے اس کے رشن داراورلڑکی کے 

ضرپست دواد وی روپ پا میں ام لا می ش ناش بپ پر لا کان وش 
موچورہوں_( والٹرا ۵م).. 
کرد بندیطرف یفن ینا کے می جازکایان 

مفققی عثائی کھت ہیں زوا میں ضر دی ہ ےک دوگواکس میں ہو اوردودفودں ا لکییں۔اس لے لفن پہ 
اح دیپ رکوس ا مر ےکم وم کا ط یک رف گان اوک یل 
ہیں( قماوییا ین ۲كض؟۰۱۰۱۰۰۲۷۹۰۳۰۴اے) 

لاس مضمترونے کے لے شرنا یضردری ہ ےراس ای اواب قد لکرنے وانے دیسلمان مدیایک مد 
وق ں کی وجودگی ای غود پا ییاب دق لیکر ےکی دوکو ان ا نک یجاب وق لکوین لی ۔ چوک ہ نون ۱ 
تاس ای یں موقی ےکر چنقصوریکردی ہواس لے وا تق ہگ .ا 














فیوضات رضویه (عِكٌم) ۱ 

دو ھت هي مو ۱ 
یل اتی مک لک نکرف سے اییاب وقول سراضیام و ذذ انڈراعلم +دارالا ما ء. جامع لوم اسلا میہہندئط کراپ 
خیبرمقلد ین کےنز دیک میگی ون لھا کے جوازکامیان ۱ 

می ایک کی سے شاد یکر نا جات موں ان ا نکادال کی اد کک شر جتا ہے اوراس وفت بس دہال جای یل 
سکنااود مس بکاایک یل برق وعترفا رمک ہ ےکی ارگ لی حا ت ا کی جا تیگ اری رع : 
پھودوس ےاجاب* بای ہیں۔ : 

یس اک ای فک می ہوںںت کیا لا مھرے لیے بی جات ہےکہ یڑک کے داد شف نکروں ا بماراڈؤ تق 
اییاب وقول ہوشلا وہ سک ےکی نے ابق فلاں یٹک پ کے لاح مس دیااورٹش نے قو لورلوں ا ولک یھی اب پر 
رای ہو سو وسر ہہت رو تی غارہوگا؟ ۔ 

الجواپب 

محر صَٰکَىلفَسومكوھی اا2 :ھک کیا 
ےکر دوج ہو( ادس میک ھیل وظیر نہ ق اس سے مقصہدحاصل ہوجا ۓےگاک مق رفا کش روط ہول اور 
اع شری طو ہوا (دا تھا کر برا یمن ہاز) 
یجاب وقبو لکی تاس ایک ہو ن ےکانچی بیان 

فقہا ما زا فکی ریاست فقبیہ کے نات شقن علا اشن شا فی علی ا رح کھت ژں- 

ایجاب وقول دوفو ںکا ای اس بیس ہونا ن اگ دونوں ای اس مس موجود تھے ایک نے ایا بکیا ٭دوہراقول 
سے پیے مکزا ہو ہاوگ ایا کا شرو کر دی جس ےک بل جال سا ہاب با ہوگا/اسباولکرابکارے 
رس ہوناجاہیے۔ 

ھردئ ےگہاٹل نے فلاٹی سے کا عکیاوردووہاں مو جودیشی ٠أ‏ ےج رکچ 2 7 
نے اپ نےکوفلا لکیاز وجحیت می دیااوردوأا مب تھاء جب نی کہائیش نے قو کیا تق دوفو ل صورقوں مل واج د ہو 





کہ یج نکواہوں کےسا سے اییاب ہوا أنجیں کےسا تقو لبھی ہوا ہو ۔ اکر اییامب کے الا ایا می کوک بیج اورٹس 
گا میں ی1س کے پاس پچیاہ اس مس قول نکیا پگ دوس ریس می شکواہو ںکواکرقو کیا ہو جا گاج بکردہ 
شرٹیس پائی جائمیں جواو یہ برکود میں شس کے پاتھخ ا بیوامردجوباحودت ہآ زاوج یا خر ذادہ ال ہیا ناباغ وص اح ہو 

























فیوضات رضویه (بلہم)ِ 


(4 
انال یتور سے یں وو رق 
شیا رد دجن بی اقاصرنے تا ضز ناک یابقو لکیا تنا نہدا۔ یل ہو یا انور یسوارجارہے ت اوراییابٰو ” 
قولی ہوا فا وا شا جار تھ ادا حالت می ہہیا ساییاب کے بعد فورآ تو لکرناش رکیل جب 
ینسح بدکی ہوا و اما نے یا وکیا ےکی لا 
2ہ وکیا۔(رفتا رکا کاب النکا ء ع7 بی ے ۸زروت) ا 


اییاب دقو لکیلج سک شر کایاں 


اباب دقول می شرط ری جک ایک بی جس می ہو اف لامش در ے بت یجن ہی ہو 
اواب کے بعدقول ماف سے این شرغبہپکردد وی سید ےا امم مشفول ہو کے 
ا لود کاب :قو لت ہوجاتاے؛ چا فاصکنای ہو فر یں ہڑع_ 

اود اگراییاب کے بہدقو لکرنے کل دا ہو جا ما فرائ ا ہو چاتاہےاورایطر را اگردو ال ےکام 
میں شخول ہوچا ایک رف عام اواب کے بقل ہوا ےت بھی عق میائ انل +دجائگا اکا 
غقرے ا۶ می پا ارک ماب ہے۔(کغخاف لقاع( .( 82/41 ) 














تشریحات مدايه 





حریات نیا والیاص لکینشی مطابقتکامیان 

علامان ہما سی علیالرس کھت ہیں ۔مصنف نے حر باتکو ایک ایال می جیا نکیا ےا لککا سیب نے وکا کال 
شری دوجو ہیں جن سے کا شرگی طورپرمبا ہواہے ۔اودفکا کی اباحت تلق متا لک یمکٹرت اورک نیل کے پچ : 
ایک الک مقام یہ میا نکیا ۔شہادت للا کے بدا لئے ا لکوبیا نکیاہے ۔ ا ں کے شہادت شرط ہے اور ش وشن 
ہش کی سےمقدم ہواکرتی ہے( اقدیر ۷ش ۳۴۲۴ء وت ) ١‏ 

محریات اح کیا لکوبتشملوں سے مقدممکرن ےکا وج بی ےک وکا اس اسباب شس سبب ددرت ےجس ے 
فا جک بات شرف کر فجناثت ہوئی ہے ۔کیوکہ تام ا کے احکام ال کے بعدابت ہوں گے جب کا کرت ےکا 

شلیل نوز ت جس ےش ری طورب رفا با ہواہے ۔ل ہا ای سبب صلی کے یی نظ رمصنف علی ال مہ نے محر انگ 

فلْيِزمرکري ے۔ ۱ ٠‏ 

ای طر ہرنل مھ رما تکابیا نکیا ہے ھالائنکی مات سے ماد دوجو رس ہیں جن سے نیا کنا حرام ہ ٹج سے ۱ 
7 ای ترام ہے نیٹ سے عاریشی طود پرترام ہے .و اسلوب سے ما نکر ےکا مققمدب: ہےکیجر مات کیاتمدابحدود اویل 
ہے جیردوکو ری جن سے اکا اباحتہمش روح ہے ا نکی تداوکش رر ہے اک ش ریت یں ال محدرددقعداوو ہیا نکردیاگیاےتاکہ 
لوگوں پر ردان ہو ے کہا ئورتقال سے کا ترام ہے اوران کے سواء یہ ہش ی ورس ہیں ان' یجن سے ا ہوڑیا حکرو 
خواوایککورت سے یا ںکرواوراگرانصا فک کھت ہو بیک وقت چا بیویاں ا نا یل رک کت ہوں 
فرق خی رمقلدین کے نز دی ک مھا ےنا کی اباحت وآ زا لکایان ۱ 

ٹل فارم نعدثا بل زدود بر طایٹس جب پیفرقہ پدا ہا شہوت پدتی یل ان او گیا چنا چان ہوں نے فی ریا 
کہ "ہت رکورت دوہے جم سک خرن شک ہواودجشچوت کے مارے داخت گڑ دی ہوادرجھ جار ]کراتے وق کرو سےلقی ہو 
(لخات الد یٹ وجدال ا ںٹیرنقلرپ 56/6) 

شحطیرک ےر زضصخب بد خن ایند ےک پیدا وگ زی خدداتی بی ےفاح 
کریکتاے(۶فاباری109) / 
فرق خی رمقلدین کن زر یک لاتدادیدیاں اش گے 

















فیرضات رضویه (باشم) 4(۰ 

اوراگر چٹ رن کین موجوٹی یی مردایک وت می چارتےزائزگورنس نیا م کس رک رو تہ لود 
ران وک اک کا شر او کھگای۔ 

(زنفرال انا 141 خرف ارز ٦1٦‏ 

اورگااودزنا ٹم فی زنک کاٹس ہوتے یا کواہش ہیں -مرف رن صاحب نے ای حدی ٹکڑگ 
ھ۶ َ8" ۱ 

اوت مس ای ان ھے ہو ےک طرئی متقام کےعلا ود فی مارک گی( سیا 
نہی۷) ای پرا ناک :اہی ال دن 0181)/ 

ہا کک نقئی دی کردرآ فی مم مح تکرنے والے پر یھی داج بی کیہ ا ںک کک دی نیل ۔(ہی 
ا'ہرلب 1گ28) 

اک او شی اد اک اکرکوک چ1 لا ای درم راف کر رٹل واج یل- 

(نزل الا مارح 411) 





نظ بازی سے جیئےکاپید ایوگ ضز أروادکھیازک سےا ا ےہاگ ر ن نول آزخےزل 


داجب ہےاودتاک(محاذاللر) صحابرکرام شی اشن پھی مض تز یکیاکرتے تے۔(عرف ارک 207)' 


ا اقم کےا کی نے دبئے رای نت نے مطالکاک اپ اصول کم لال انئش سے ہر کی یل مم 


کوص رنآ یت زیر مار میٹ انکر ادلوکوں ےکک کیا فرق دہاش سے تی ککلٹیں 
ریچ یو یک دمحا فکریں شافاد کاڈ اپ ایق رآن دحدیث ے ایپ رکا لے بجاۓ 
ُا رن وعدی ‏ کرنے ےد رو ڑا الا نا چعلار ےا یت پان گرد ر1 لن وحدی ٹ کا متطالبرکرۓے 


تھے ءاپنے انی عاص کے ذر یی کوام شی دی بات پیلد لکن مہب ش لپھی اور دن ران ےا ان ہے ا لک ۱ 


جواب یل احاف نے جو پیا نکیا اک کو مآندپسو رھ کور ہیں۔ 
حریات ابد ےکا ںکیاقزمت مم غیرمقلد نکانڈ نی راختزائ 


اش اب نے اپنےاخت را پیل اھ نات ابد ےا کرت روص ہابت یگل 


سککخلاف امام وکا فی لا طف ایے ال کے بدائول ساب نے ری ٹن یکیا۔ 
ایر اگرخ ات ابدیے یا حکر نے این ہن ہما وی او خال ےا کر او گرا سے ا گی 
کر لیا موی رمت وش لہ سیقول کم لاق اکا مد ہے پا دی جا ایکاٹ پترام ے۔ 
( وی تاشی خان جلر ص(468) 


ووٌُُمبو ےمان 





















فیرضات رضویه (طلا) رہ 
.- یھ ہیں اس الا مکی قیقت؟ ِ : 
ال سے پک۴ ماف کی دضاح تکری ںآ پ جعفرات ایک بات یکھلی نک ری لن فوعی تک ہے ...جن کے 
لئے قجرسے پر ربجلد ہف گی ہے ۔اس لے مکش کی گ ےکآ سان الف ظ میں ا سکی دشا تک یفن ان سے 
اھ دای ھا اب نک یبدا ے قو ان را ا مکرنے سےبہتر جکروہسوا لکرس ےھ بے 

سب سکیل اتاد کت کے ذ رڈ ناکرا تراغ رف لک نے کے بودا کی حدشش ص رت کے جوا ےیل 
کرنا لین می نے وأف کی ںکی۔ را ا 
حریاتاہد یی ے :کاب مم فی کے مطا لق مزآکا بن ۱ 

٠‏ ایی رمقلدین کیم کڈ ہ ےک ٹھاوی جلد وص 3 تزمش دا ود یی موجدہ ےس تی ماں ے ہیا کو 
سے ترما سو ںکرا نےتا مکعطا مھا ہز ال پرا رر اوک مزا نافذ ہوگی اور یسر فمقیائ کے ناف ہو جہاۓ 
گا کے لے ماشرت شش اوراگرای نے ڈیا تا چےکرکیاماشیت دڈ کی صورت نی عدنف ہوگ ی طر 
حر سے بلا ا کت2 بھی عدنفہوگی۔ بی اما موی اث لاو مان ری رتا عل یکا ہب ے- 

خورفر ماپ ےک رای مست کی تن صو رج ہیں 

(یل) ریت ہم ےی کک اما کیا گرلال اد ائ ےکی کفرد رق ہوگیاہے اس پارڈ ار ۱ 
شرکی سزانا نز ہوگی (اور رف عمقنا ای سے نافز بویا ھی مباشرن ریس او اگرترام و چائ یوک (صرف نیا حکیا 
شا ام باشرت نگ ) کیا تا کے لے شرماکوئی عدادرسزامقر نی ے(الہت ےکا ررگا) 

(دوم) ٹلا کے بعداگرای نے وی دماشر تج کل ریذن ہے .ابق اس پزہ' گی حجار ہوگی۔(سععم) افروح 
کے اگ کین ریات یی ےکی کےساتھزح اکرلیاق اس یھی ز نکی حدجاری ہوگی- ۱ 

ا ا کہ کیا ای علی ڈیم نے یش کے لے یک زا ام دیا جوا کے بارے یں خی مقلد من 
کے۱م) وی شوکاٰ فرات ہی کہا نے یل را مکوعلال ھا جک رکےلدز رات جس سے ہے اس لے کیاکی زخل 
الادطارع ۹22:7 )٥یا‏ کی مزا نیش بہار اوکی ‏ زا ی- 

ام حافط ئن الہمام ھی رحتتاللرعلیفراتے ہی کہ راگ یک مزا بلارسیاست وت تی (ئے فی (8د 1اس ے 
صافظاہرحکماخا ڈگ کیہ زئاس ہیاس می کہ کس زاحدے باتزی* : 

ان ڈیکود ەستل تر نے ا رح پی کیا شس سےگاہہود ا ےکماموطیہ تعجر مات ابی ىے اکا 
کاٹ لی میمت ے ایارک ہیں اورقرآآن دحدییٹ سےص رن سی الف ہیں (مواؤاوز ٢)‏ 

ڈدرافورفرمائی سک یرمقلدی نکا ٹل :لودھائی مسلمان کے سان ای ما کو یں یٹ کر کیا امٹفارکنتاپسوائۓ جس 








س. آجحیںیںںں۔ى۔,ِو 


بی 
۱ 
۱ 
۱ 
7 





فیوضات رضویه (لمم) ٠‏ 





کک مقلد بن ضر ےک ےا ا 

یلا طظظر ای وق یکو سے بات دی سے شا فی جات :درقار(جلد ام 179 بای ہے 
تق ز اق یکیا ا ےگا اگ جلد 2 148) مم کرات رتاک زادگ جا ےگ 

لھادی( لد مل  )97‏ ہےکسسیڈناے باگنادے ولکن یجب فیہ النعزیر والعقویة البلیغة ا لزا 
تخت تین ہزاواجب ے-_ 

سم سس یر سرن سی ھساڈ 
ے(ّاقدیت 5( 42( غحاریح 2ص(6و) 

۴ اسے مراق با لوا زا کر بر ہے پلگتقیقتٰ بی ےکی رمقلد جوم جودودور کے ہیں ا نکیتحریف یٹ ٠‏ 
ہی تل نمو دویرظلرے۔ 
ماں اورداد کی طرف تنحم تکایان 
.مان طلا تس ال ان 5رڑع ہاو رکبکئو ین 3 پر مود 

تعالی َِحْرِمَ عَلَکُم أتيَنكُمْ وََتَنكُمٰ4 وَالْجَدا ٍ 

۲ َزْقَِثْ : وت 
رم ۱ 
زرییکیررے 0" پل دادیں' 
انیوں کےا شادیکرے۔خواودومردو ںکیطرف سے ہوں با خواط نکی طرف سے ہوںا کی دیل اتا کابیفران 
ےد تر ہار ناویا را قردد یں اہ سو می شال ہو گی 4 ئ2 
کک ں۔باجرا نک ہمتت'اجھاع'کےذرہیے غاب ت ہوگی۔ 
ت.- رش نکی 0٣یھْ)‏ نے حم ت انی کےعو رپ ہیا نحگرداے 








7 
۹ 
5 
جم 
2 
0 
1 


راتا کاٹ لکایات 


میں می ؛پچو پھیاںءفالاکیی ھت ہیں اورپ انیاں ہیں سان ےئار حووت ا 


گل ر ناداٹھما رام ے۔ 
٦‏ او ش ددل پداد ال نا ےگا پک ھا او ا ۰ 














فیورضات رضویه (جِلٹم) : ان4 تشریعات مدایه 
۴ پٹ ا کی پا یا کا لبون راودا سے ید ہک سب بٹیاں ئل یں- . 

۳ بن ا لک تی من (مگی علائی مجن (ہا پکی شرف سے گی شال بن (ہا کی طرف سےسو تین رائل 
ودای رپ پھئی ول اود ینلم اس کے تچ در ہ ےک یبھی ول ہیں 











1ئ حَرمَهٌتُسْزْص عَلْكَ فی 
اث وَالْحَالات الْمْتفَرَفَاكُ وَبنَاث الإخوَة 


المتَفَرْقَينَ لن جھَةالام عَائَة ‏ 
رق 


. ٠ف‏ یں دیلو ں اھ ( درا چاو ہے اک لآ اعد کے در 


پٹ دی یو کس اتی( شاو یکن جائزں ہے )اگ چددہ یچ کے لی کم لق ہوں اودا کی ول زس ٠۶‏ 
ساپ ان کے۔اتھ اف یں کے سا او ےر اذ پچ وی کے سا خالہ کے ساتھ(شار کن ہانونیں ہے ) 
ینان سک مت نمی سد ےا یت ہے ا مق رک پیا شال ہیکت 
خی ای شال ہو کو یھچا ںیشال ہو کا دنم کت ںی شال ہیک وی و 
جہتعام ے۔ ۱ ٍ 
رما تکوئع اکر لن ےکاحمت مل احادیٹ ٰ 
( حعیت الہ ہیر کچ ہی ںکہ وو لکری ماد عل لم نے فر ا ا اود ت کرای پچ یھی کے ساتھ اپ ار 


























فیوضات رضویه (لٹم) (4۵۳ تشریحات هدايه 
ھا چا ادرشکائودت وا لک خال کے ادا تام رھاہے_ , ×- 
( جعاریم) کو شریف :ملسم :مد ینئر ہی 
یی ادرخالہےصوعیت مراد ہے خوش ھی اود خالہہوں جیے ااکوزت کے پاپ اوریا کا نیا چازی 
ہوں جس ے ارت کے داداادر پا ذادای ال س ےاو کے در کی بن اورن یڑ ال بای سے ادرک د کی بن ۔حدیوٹ شض 
پچ یھی بھی او الہ پان یک یھ انقاقی ےکیٹ نے اع دقول جا کے بارے میس کپ چا ہگااس لے یکر مکی 
علیہ لم نے صرف انی ددکا کر ہفرایادر ان دنو کےعلادواویھی پھےگورٹس مکی ہیں ج نکوبیک وقت اپنے تلاح ٹل 
رکناتام ہے : ‌ 
۔(٢)‏ صفرت اب رر کیچ ہی سکرو لکرن سی ان علیہ یم نے ا ےئ فر مایا ےکی عورت سے ا لکا وی کی 
سو ودکی ٹا یاکورت سےا کیک مو جورم پا کیا جائے ادرال یئن ذرا با ےکس یاکورت سےا ک خال 
کا سوجھدگی یش یا اقودت سےا لک پاٹ یکم جدگی می کا ںکیاجاے نآ پل اطلی رم ےرا ک) پڑےرشر 
وا یی مو جودکی ٹل اد ٹے رشنروالی سے او وی رشتہوال کی موجودگی می ببڑی رشتوالی سے اکا ع کیا جاے ( ت نرک الودا ور 
داد ضمائی) اوسائی نے ان رواب ےکر بنبت اھتھاک کن لکیاہے۔(سعگوۃشریف :طلدسوم:حدی ےلم 3894) 
عدیثکا جس راجزرلتن (لاتنکح الصغری علی الکیری ) ار درام حدی١ٹ‏ کے پیل جزم”ی(ان تتکح المرأۃ 
علی عمتھا ) 7 کے مکی کید کےےیطو رپ ہے چنا نچریڑےرشہوالی سے بھی اورخالرراد ہیں او چو نے رشدوالی ”گی 
اور بھانگی مرادرے ۱ ٦‏ : ٰ 
۱ (۳) حفرت اہ ہریرہ شی رن سے ردایت ہ ےک رسو لک مال علیہ دا لہ یلم نے ارشادف ایام لو کی یی 
اور بھاٹھی خاکوایک شف کے) ڈیا یش اکٹھانرکیاکرو۔( سفن ضمائی:جلددم:عد ینلم 1201). 
(۳) حطرت اب یرد شی الد سے ددایت ‏ ےکہرسو لک ری مملی ال علیہ دلہ یلم نے پھوچھی کے لیا میں ر نے 
ہدئے گی سے کا عکڈڑن فرب باادر ال کنیا شر بے ہے بھا نی ناک فر بای 
(۸)حنرت اب یرد رتافد ددایت سو لکرک مل لعل دالہ لم نے ا ف ایا اتوس کےئامش 
کر ےکو(ایک )کی یکو یھی کے ساتھ اود دص رے ) بھاٹ کالہ کے را ادا انس یی یھی خی 
بای کے اھ کرت ےک (خن ضا :جلدوم : عد یٹ ر۴۰۴۵) : 
محرما تل افوا کی وضاحتکایان - 
لی ءرضائی اورسسرالی رش سے جوٹوٹں مردیپترام ہیں ا کا ما نآ کرٹ ہو رپ ہے :معقررت این اس فرماتے 
سار تہگور٘یں بو رنب بترام ہیں اورسات وس لی کے پھر پ نے اہ ی تک حلاد تکی یس می کو نکیل کیو جک ہی 


- 








-__ ستم 


فیوضات رضویه جلا) ٠٠‏ تشریحات عدایه ا 
رش ںکاذکر ہے جپورعلا ارام نےۃ متدے!اس لا لیاے : 

چفرات ےک را ہی اترام ےا شرع رضائی ما ںگگھام ے بفارگ 0-0 
بھی ا ےرا مکرلی ہے جے ولا دتکتاممک رج س۱ل یس ہے رضاعت گیا دوترام ہے جونسب سے ہے بی تہ نے 
ا ہش ہے پا یصو پھض نے چو رت نو کی ہیں جوا کا رک فرد ں گکتابوں نی ذکود ہی اکن تق بات بی کال 
میس سے بھی فسوی نویس اس لئے کسی کے پ مض سورس ضیدت مج بھی پائی لی ؤسں اوران نصورقل میں ےق صرف 
مسرلی رشنکی وج ےترام ہو ںلہزاحد یت پراحترا مار از چٹ ے_ 
سرت سے 

با سک می سے خر جا جیپ ےکیاارسول انی اڈ عل مآ سر میرک ما ؛وسفیا نکال کزو سے یا عک 
جے۔آپنےفرااک 7 رت جآ پکوعال٭ یں نچ ریس اس چھلا کی بیس اپنی نکی 
کیوں شال لکروں؟ آپ نے فرمایاا نکی دہ جوا سم سے ہے؟ کھاہاں ۔فرمایا قددہ ٹج زا وع ےترام ہ ےگوہ 
2 اریہ ہے جوفیرےاں رد پا ہے دوصسری کہ اگراییا نہ ہوت بھی وہ بے پیتر امیس اس سل ےگوہ میرے دودر 
شریک بھائ یکا بن می رکا فی ہیں۔ شھ اوران کے باپ اوس کڈ نے دودے ایا سے دای ںاما ینس مھ پر 
7س 

ارگ کی رایت ہے پہالفاغ ہی ںکراگرمی را ما ام سم سے ن ہوا تا تی دو ٹھ پرطا ٗی ہش اصرف میا حکوآپ 
نے حم تکااصص لق اردیا می جرب چاروں اماسوں سان فچیہوں او جو رسلف وخل فکا ہےہ می اک ہاگیا ےک اگردواس کے 
پل پر یرہ وش پاتی ب2 ھی ترام ہے ور ننکیل ٠‏ 

صحضرت ما لک بن او دن حدالن فرماتے یں میرک بیو اولا مو 0528ە8ۃء7ء8ء ۰ 
مو تک شھے بڑاصد مہ ہوا تی سے مب رکی انتا تی لا قات ہوئی 19 آپ نے شجھےمغموم اکر ددیاق تک یاکرکیابات ہے؟ ئل 
نے واقدسنای 2ۃ آپ نے فرایا تو سے پھلے خاوند ےکی ا کیاکی اود ےہ یل ن ےکھا ہا یک کیا ہے او وہ طائکف یل 
رتقی ہےفر مایا ئگراس ے نیا حکرلویٹ نے ق رآ نکی مکی یتپ یکچ را کا اکیامطلب ہوگا؟ آپ نے فرمایا یلال وقت 
ہے چک ای نے تیرے ہال پر دش پا ہدادر د ویو ل تار ے طائف مھ وق ہے تیرے پا بے ای کا کی انام ے 
جن یقلباگل بے ۱ ۱ 

ححفرت امام مال ککابھی ول تا پا :این تم نےبی ام یکواختیارکیاےء ا ےش عافد یبدانڈنی نے ہم ےکہا 
شی نے می بات این تی کے سان بی لی تپ نے اے بہت شک سو ںکیا دق تف فرمایاوائل عم ہت ر سے مراویم 








ہ ےی ےکتعترت الوعبیدہ سے مردئی ےکہ ہاں جوکنٹرکیت ٹس ہداوراس کے س ات ھا لکیل کی ہو اس کے پاد بے میس تر تگر 


ھی 


































فیوضات رضویه (طلنا) ے4 تشریحات مدايه 


کے ول ہو ایک کےےبعدد سرک جا ہوک یا2۳ آپ نف ااۓ پن سک ا سکیس تق 
ریت اص پ نے ای ےی ال کے جواب ‏ ف مایا ایک یت سے پیطال لوم ہولی دوس رآ یت ےتنام 
ا ارت َال یہد ٰاۓ ج ںکھناءٗ شا یکذ اضر یکسا زن کی 
ارت سے چا کٹ ےگا ای تک :وٹ یکر ےا لٹ اتی نے اے ایاج می بھی حر قر اید ےدیاے 
یت ماحظہبواورفلاء کے دی ک لیت ام اح ےتا پگ ر جوردای ت رت راو رت این عال گا جال ے 
لن تسگا ودان الین ےو بی اس تلق ہیں 7 : ۱ 
مت اقادوفاتے یں یہک لگا وگ یکیاڑگی ا طر ہن قد ری یرش چلا جا سب اترام ہیں تال 
علیہ گال رت یرایت دورد جآیت (ذخصلدم بھن) سے مرا رت ناما رف را ہیں ان ےئا 
کرناے و : 
رت عطا فرماتے می کہ ذو رشن کررۓے جائی کپراہٹادیا جائے چھیٹرہو جائے اورارادے سے مد یھ جا ئے این 
نے سوا لکیاک راگ کا ودت حی ک ےگ ری ہداوڈر یں یہاں دفو ں کا ماک ہی ایاگ وکیا کیل اس 
پمام ہوئی۔ 
ماما جرف مات ہی ںکریصرفخلوتاورتھائیہوجانے ے١‏ کال یک مم تاب تی ہو اگرمباشر تکرنے اور 
. اد لانے سے اد شگووت سے اس کےکضمویطرف د بے سے پ یا لاق دے دکی ہت تام کے اما سے یہ بات خاہت 
ہو کیک ام پر رام نہ+وگ ا شیکہ جا ہوا ور بای تھا بی ںکھ یتر رام ہیں جقہا ریا دایدیال ہیں 
نی نے الک او ںک وا امیس ہاں گا ےکا ید فا بہواپسریتزام ہج اوریگہ جآ یت(فلما قضی 
زید منھا وطرا زوجنکھا لکیلا یکون علی المومنین حرج فی ازواج !دعیائھم اش از نے کل سے اپ 
حاشت پورگ کلت ہم نے اے تیر ےکا میس دے ذ یا اکہوینول پرالن کے نے پک ڑکو کا ید لوں کے جار نے می ںکوئی 
یر ہے :تفریت عطا عہفرماتے میں اچم سنا اکرتے ےجب آ تضریے“ لیانشعلی کیم نے حعخرت ز یدگ بے نیا نکر 
.. لا کہ کےۂشرکوں نے کسی ںای شر اکر دک ا پآ یتبادرآیج(وما جعل ادعیاء کم ابناء کم) اورآیت(ما 
کان سحصمد ابسا احمد من رجالکہم) نازل ہوئی یی بینک سیل ےک میدگ تام ہے رتہارے لے پلک لڑ ےرتا 
ای اولا دک ےگ می ہیں1 تحضر تلالع لم می ےی مرک با نل ٠‏ 
جن بنئفرماتے ہی ںکہ یآ تہ ہیں بی تما ےلاکو ںک وید ال تہایی سای رحضرت طا و ابر کی مز ہرک اور 
ول بھی اسی رح مردکی ہے می رے شال مم ٗجم سے مرادعام ہیں لق ول پہاادرشی ررخول دونوں اتال میں اور 
تصرف نیا نکر تے بح یحرمت نا بت ہو جا ہے۔خوالحیت ہوئی ہو اہی ہوایں معلہبرانقاقی ہےاکرکوک یش سوا یکر ےکم 











فیوضات رضویە (جممث) 

رض ئی ےکی مم تکس فابت و یکیونگآ یت یں می ین ےکاؤکر ہجو جواب یہ ہ ےک مت حض لی لعل ےم 
کیا ای حدبیث سے ثابت ہ ےکآ پ نے فرمابارضاعت سے دوترام ہے جلبت سےترام ہے 
رضائی بی کی بیوئ کاحصت پراہما ںکایان ۱ 

مرکا خمہب میا ہ ےکددضاگیا ٹ ےک یئ بھی تام ٹج لوگیں نے تاس پاھاں نق کیا ہے۔ گلرفراتا ہے دو 
بنوںکا یا یئ کرنابھ یتم پرترام ہے ای طرح می تک لوڈیوںکاعم ہےکردوبہنوں سےایک دی وت وی ترام گر 
جا لیت کےزمانہ بی جوہو اس سے ہم درگز رکرتے ہیں لی معلوم ہواکراب ریکا مآ عوسی وقت جا نویل سے اوریجگہ سے 
آیت(لا سذوقون فویھا الموت الا الأقَةالاولی "اذ امو ت مآ ۓےگی ہا کی موت جوا لی سوہ یت معلوم 
مواگہرا بآ موی موریتں1 ے گی ۱ 
ساس اورسو مکی ٹیک یحم تکابیان 

َال تام مرکیہ َّٛى تَعَل یه از لم يَذحُلک بترل لی (وائیاٹ یمیکم)4 

بن عَیْر قد الأحْوْلِ رايت امرآیہ الّیْ ةَخَلَ ها4 لسْرّتِ قد الذْْزْلِ اض 


فسَوَاءً انث فی ججرہ از فی جج عَيْر4 ٤‏ ذِكر الیعجر عَرَع مَعْرَجِ المَاکوَلا 


تمہ : ۱ 
فرمای:ادد ہی انی اس یئک ماں کے ساتھ(شادیکرنا ات ہے )جس آاں ) کی بن کےساتھااس نے دفخو کیا ہیا 
ول نکیا ۴داس نکی دی لال تھا یکابیفر ان ہے:'ا یہار بیدیو ںک میں اس می ”ٹول کی قیونیس ہے۔اورضی اہن 
ا ید یکی بٹی کےساتھ انز ہے جس کےساتھواس نے دخو لکیاءکیوگ دخو لک قی لم “کے ذر یج مات ہے خواہوولڑی 
اس کے پرورش ہو ای در ےکی زم پر دش و کیونکہزمیپردش ہونے کاذکرعا حاددے کی نف رکیاگیا ہے۔شمرط کے 
ود کیاکی ےی وب ہے :علال ترارد ناک مقام پردخو لکائ اکنائکیاگیاے- : 
سا کی حرمت دع یل اسلاف ےروایات 
طوَأَمَيَث سس اگ پکرخر اتا ےسا مرام ےجس لٹڑکی سےنکاح ہوا ہج دا ہونے کےسجب اق کی ما الپ 
“ تام ہوگئیخواوصحب تککرے یا کرےءہاں شس قورت کے سات کا کرت ہے اورا ںکیٹڑکی ا کے ا لیے اد سےا کے 
ساتھ ےت اراس سے عحب تک تو ولک رام ہوگی اگرجبامعت سے پل دی ا کور تکوطلاقی دے دک فو ولک ال پرترا یل ء 


یھ" لی 

















فیوضات رضویه (ملاشم) 
ای ےا لآ یت می پرقید کیپ لوگوں ن تھی رکوس اس اودا کی پروی شکی ہوک کیوں دوفو کی طرف اد ٹیا دو کچ 
ہی ںکہا ا لچگی ال وقت رام ہوئی ہے جب ا لکالڑکی سےا کے دارادنے لو کی ور زنیٹس بصر ف قد سے تا عورتکی 
اترام ہولی ہے نود تک بی عفر تم فرباتے ہی ںکہجی رٹ نےمی کی ے متا عکیابچردخول سے پیلےحی طلاقی دے ‏ 
دا دو ا کی با ےا حکرکتا ہے جی ےکہدی یل ڑکی ےا سک ما ںکوا یطر حعکی طلاق د نے کے بحداحکرسکماے- 
تفریت زین خابت سےپھی لی تقول ہےایک اذرردایت ش بھی آپ سے مروکی ہے پ فرماتے تھے جب دوکورت 
می رد لیم رجا اورہییفاونداا کی مرات نے لے برا کی ما ںکولا حر دہ ہے پا اگ دخولی سے یلا تی دے دکی ا 
گرا پا ںگرگکاے 
رت الک نک نات ہی ںکیرائ ایر رے باپ نے طائ فک ایک عورت س کرای بھی میس ہوک یکر 
انل کا با پ مبراچچافت ہوگیاا لک بیو ]شف می ری ساس ہیدہ ہوئی دو کرت مالدانن میرے باپ نے جھتی شور ہد کال ڑگ یکو 
جچڈڑ دو اورال کی مال سےا حکروں میں نے حترت امن عاس سے میلو چھا 2آ پ نے فرمایاتمہارے لئے ىہ ات سے 
میس نے ححضرت ائین مر سے پبچھا ق انہوں نے فرمایا رہ چائزنیں نیل نے اہین واللد سے ذک کیا ان ہوں نے تو امی رممادبیگودی ۱ 
سوا لکیا حخرت ای رمعادیہ ٹ تفر با یاکریش تق حر ام وا لکروں ضرا لکرعرا ق چان او رکا حعالت دسر ہے ہو 
معاللہ کےتھام پہلوتمہاری گا ہیں کے سان ہیں .ورس اس کے علاد بھی بہت ہیں ۔ نٹ شداجات دک نہانکارکیا اچ 
مہرے ہاپ نے ایناخیال ا لک ما ںکاطرف سے جالیا- 
حفیتعبدائل ین ذ بیرف ماتے ہی ںکرگور تکالڑکی اورگود تک ما کا عم ایک دی ہےاگرگورت سے دخول نکیا ہو 
دوفول علال یں بن ا کی اسنا دہج راوی ہے بحرت یا ابی ول ےپ تیراو رت بن ا گیا یرف 
مئے ہیں 
حر ءواوزینے اس ہیقف فراا پیشوا اح ہے اپوائن ام بن گھ بن صا 0 می م دی سے 
صقر ت الکن ودای ک ےت مر : ا و 5 نے اپے ار بقوی ےجو غکرلیا ین ان می ےق 
فزاروکی شراخ قبیل مور کے نے أیگگورت سے مکاح کیا چا کا یذمال ین پرفر یف ہوا حفرت ایں سور ۱ 
سے مل ہپ چھاک کیج ا لک ماں ے کا کرنا جا کن ہ ےآ پ نے فر ایا چنا چا نے ا لک یکوطلاق دےکرال کال 
سے کا ںکرلااس سے اولا یی ہوگی ور ضرت ان سحودد یتآ ئے اوراس مکی کی تذ معلوم ہوانکہ علال نویس چنانچھ 
آ پ دای لکن گے اوراس کہ اکا ل گور تکوا لی گکردے ہیھ پبقرام ہے اک نے ار رر ا ن گی کی اوراے! گ/دیا 
جہدرعلما نی طرف ہیں لی نو صر ف عمق مکاح سےا مین ہونی جا وہ ا کی ما سے مباشرتہ کی بو ہا مال صرف 
لڑکی کےعقرکاب ہو تے کی ماع موبالٴ ہ ےگوماشرت ن ہجوت ہو 











فیورضات رضویه (ِممٌ) 
زف ریا یہی رو کی ہوک ووٹرکیاں جوتہاریکود می ہوں د ایم پرترام ہیں بش رطیک تم نے الن سو بی کیو کی 
مار عحب تک ہوجمپودکاخر بل ہ ےک خویش ہی ہو حرام ہیں نیدب اییالڑکیاں انی ماں کے ساتدقی ہولی ہیں اور ١‏ 
اپنے سو یل او کے ا پر دش پالی یں ا ےیک گیاہے کول فی یج آیت یش امت ولا تکردر:-- 
فعیاتکم علی الیغاء ان اردن تحصنا ) تاریو یں اکر پاککد ام رہناچا ہتقی ہوں تو تم ایس بدکادگایر پاشکرو 
ہا لگا یق دک راگردہ ناجنا جا یں صرف ا قبار داع کےغل کے ہے نی کر گر و خودایی نہ ہو تی بدکاری یر * 
فا ہرد ایر ا آ یت شی ہے کوٹ اہ :ہو پج نج ترام عی ہیں.۔(ای نکی ر) 
ایگ کی بی سے کا کیگمانمت 
رت کرد شیب اپ دالرسے اورد وا داداجطرت راڈ سر تت ہی کرو لکری مم اش علیہ نے 
ف رہوش عورت سے نا کرے اور ا سے جما کر ےق اک کے لے انل ہو کا بی سے جوا کے یی شو ہر سے 
ے) اکنا جائزیں ہے بش رطی ہا بیو یکوطلاقی دے چک ہد یادہم ری کہا ید گکواودا کیٹ یکوایک ساتھ اے 
ار رکتا ا صورت می بھی جائونٹیں ہے ) او پٹ نے شس یعورت نے ٹیا رقاب ال کے لے ابا تو 
کی ماں یش اتی ساس سے کا کن انیس ہوگاخواہ اپٹی ئل منکوعہ سے جما کیا ہو یا ادا گیا ہوسا رد تگا ارذ 
نات کا ہے او رکا ہ ےک یبد یٹ اپقی سد کےا ار ے یں ےک یمام رت سید 
ٹف سکیاہے اوردوددفول حد یٹ روایتکر نے کے ملسم سعی شا ر سے جاتے میں" 
اکر بعد یٹ اپ راویول ےاعقبارےل ند ہیں ین اپپ مد وی سار ےتا 002020 
جلموم عیا نکیاگیاہے ددق رآ نکی1 بت کے ماق 
عدیٹ شلاپ بیو کی ٹی سے اکا کے عدم جوا زکا جویم جیا نکیا گاج دوق رآ نکر مکی ا لآ یت سے خابت ہے 
چنانفرایاکہ اورمام ہی تم پتہاری یو یں کی دہ یٹیاں جو ان کے لے پیل شو ہر سے یں او تہارک پر وش یل ہیں اور چھ 
تمہاریاان بیو یوں سے ہیں جن ےت فا کے ہورکم ےن یولوں ے: بماناگیں کیاجتر ال مم کو یکناپی ں رم 
١‏ ان کی میٹیوں سے کا حگکرو ساد یی ںیقی سا سےا کے عدم جوا کم یا نکیاگیاہے ددت رآ نکر کی 
لق آ یت ےنات ہے۔ اودتمام میقم ہا جیلو کی اگیں۔ ٠‏ 
لاف زی کلواطتس بترم تطاے 
ہیگتیگیقائل ذکہ ےک اسلام ای افراکے لے ج ن زاون کا ال ہے ان ٹس سے ایک یرہ ےکمہفائل فو لکی ب ن٠‏ 
اں اددجٹی اترام ہنا ر6 ماں پپ وا ار ا کے لے می کے لیے ما ای یں 




















[ فیرضات رضرید(ہلگ) فی4 تشریعاتمدليه ] 
(تیگوں,خغ1ل۹۷) 
اج ا ارت ےمعلوم وا کر جیا ےنا انار ود تتھ ورک لیے بی ادرف وک ریب 


اکر کے ذریے امتدلا لک لیت یں ۔اوراس کے بد یی ہز یک ابا تع غی رہ سے لاتے ہو الام فق رم 
کرذپے ڑیا۔ 


خاش اد شال شڈ .الام ےےمماہرتن ئل ارت :ول ۔(ردلمحتار ‏ کتاب لکم) 
پا داداکی لو ںگاتمتکایان 
کال دبا رین اد0 لق نال (را تراما نَكُع الزکُین : 
. اليْشاع) لرَلابائْرا نیہ زکی أرلاوہ4 بِفَرْ ال طڑحاقزل اکم بر بن 
ایگ4 وَ٤َگرَ‏ الَصْ>اِلاسْفًاؤ ات ابی یلا نعل ان 
صاقو _ 





لم 

ربا دق اپے ا پک اپ اہداشی ےلیکا دن کے تھ(شاد کر جائڑے )ا کا نل اتا کے 
ران !دق ان کک راھدا جن خوش ن کے رات ہار ا باڈاہداانے ا کیا2" ساووندگی اپ ےگ وو 
ےم اھ ولاک ال۴ ےسیک بد کے اتھ(شاد کر جائے)۔ا کید ل تال ا فران ہے "اور 
تار ےکی یو کبیا 'یہاں نع کرای ےکی گیا پت ازم نے ٹے کات ہونےکوس اق راردیاجان ےا 
ل الا یرب یں شا ال بوکرعا ل قراردگیاے۔ 

را بکارمت رف این 

زلا زا ما نع بک تنا اما ذسلت کا نأ ره نام“ 

تَا ۔)(الیساء:۲۲) 

اپ ددگ نو ےائ 7 رکز اود نک بمل او بک ا وو 

(کزلامان) 

1 تسکش یف ارت اتکی عدے رد ہےکردول اڈ الہ )) 
مخ رت نے فو ینک مات کل پل رش :شقلٰ کے اپ لن حا یکیانے :نا کے بعدا تال 





/ 





: 








فیوضات رضویة (ثم) . 
سی مو ںک توم ت میا ف راہ اوران کیاشظی ماود تیر ہکرت ہے یبا ت کک باپ نے سیاثورت سےصرف ہکا عکیاای 
دو رفصت ہوک یگ ہیں1 لاق ہوک اپ مرکیافیر: بی دوسبپ اود براراستہ دی رآ یُت(ولا تقسریرا 
الفواحش) ار ائیواا نٹ کام سقری بک اید نکی ا رونا پشددہواورفبان ےآ یت(ولا 
شقسبوا اللزضا :زا لکےقریب ض جا ؤ یقن کام اود رکا رادہے یہال مزیدڈر ایا اکر یکا ہیفخ ل۷ ا جال 
خفم ہبی بڈاراامر اس سے باپ بے مم عدادت پٹ چائی ہے اور رض قائم ہوجالٰ ے٠‏ 

می مشاہہ یس7 نا 0 ۲ 1 
یا رکتا ےی وج ےکآ تیر تس الش علیہ کی دی امات اشن تا ند ےکی اوداصت پیش ماں کےت را میں 
ود یش می ًل مک یدیاں ہیں اور پ نل باپ کے ہیںء جگہاتاعاثابت ہ کپ کےتقوقی یاپ دادا کے تقزق 

: ےگگیا کہت زیادہاود بہت بڑے ہیں بل پک عبت خودانی جانو ںکی عبت برکھی مقرم ےصلدات ادف زدسلا علیہ ریگ کہ گیا 
سےکہیکا مال اف کا وجب پا دمادات ساب جا کا مکرے دود ین سے مر ہا ےگیکردیا چا الک۷ 
. لی :یت الما مٹش بطورنے کے داخ لک رلیاجائۓ ٠‏ 
من اورمسنداج یں مردئی ہ ےک ایک مھا یکو رسول ا رسکی اشر لی لم نے اہن کی طر ف کیا مض چناپ 
5 بیوکاسے باپ کے بعدناں اتا اکا یک رڈالواددا کے مال پرچٹیراو : 
ٰ خقزرت برا ءبن ما بفر مات ہی ںمکرٹیرے چیا اث بن گی را ات ن ری سی لعل دک مکااہواسچنڈ نے 
میرے پا ےگ رے مم نے پچھاکہ چا حضورسلی ال علیہ یلم ن ےآ پکوکہاں یاہے؟ فربایا انح کی طرف جس نے 
اسپنے با پک دک سے نا ئکیاہے جھےگم ہکا کاگردن ارول (مندراص) 
محکوضراب ہے گا حکرنے وا ےی گیلایان 

اردباس ارک واج ایا ا از 
الغا کے اجھ ی ایک نشان تھا نے الن سے ٹوچ اک"آ پکہال جار ہے می ںخذنہوں ےک ا ای یھی نے ان بکاوی 
سے لکاں را سو لکری سی لعل لم نے بارش کے با یپا کہم ا کام رکا کر پکاخدمتش 
ےا ہںب(تزگل) امو ایک ادردات یس سمل ابع ماود دای ردایت می یو کال رد ےکپاک 
تحضرت یل اش علیہ لی یلم نے تھے دا ےکی ا سکیگردن ماردوں اوران ککامالی واسیاب نے لٹ اورا رواےے ٹل 
میرے امو ںک مج میرے پا یا افظ یں لا شف ہیکت دن یاز مت بای عازب کے 
ماسول تھ بابچاتے؟ أ 

کر وٹ ۰ت 











کےعلال ون ےکا ید در تھے دم کہ 





فیرضات رضویه (جلٹم) 





ات می ابو رشان ایک جنٹرارے دی تا کر مق گر جان بی یک وک کاٹ 
لود ۴ لئ در باردسا لت فرتاددے۔ : 
علا ری شا یکتے ہی ںی قحضرے یت رت 28 






کی دی ےئا کر وٹ پیخا مل ایارک فوف دک 7 ین سکیی با سکا یتید ولگ تھاکہ با پک جوا 
کے ات ا کر علالی ہت اکر ایت ش از یا عقید و کت تا بذا اس شر اید کش ۶۷م 





جانا ےاورا بت سو لکر لور کال داسیاب:ض گر مر لیناجائزدے۔ 
نی ماں سے نکاح حرمت ب اما 
اس برا علا ءا اجمارح ےکم مج گورتدسے باپ نے مباظرت 0 08 
عوزت بے پوترام سےء اس کر جما من ہوا ہو تصرف ماپ شرت ہوکی ہو یادواخعضا رد کے ہوں جن ن لازنا او شی ہو ےک ضورت 
میں خلال نیتھا و اس مس اخلافژے۔ 7 و 
٤‏ امام ارب اس صوزت می بھی ال بر تگال کے پرترام جاتے ہیں : عفان مک کے ا واقعہ ےبھی ال دای تک 
تد لن ہوقی سےکحفزت زی نے جوحضرت مداوہ کے موی تھے حضرت معادیر کے لی ایک نی خر یی جککرے 





۱ رن ککی ادرف بصور تی اسے بر جن کے ا اید یاان کے ات یآ ایک ٹچٹریی اس سے اشار ءک کے نے گے الع تھا : 
"اگ یں ہوتی رک گے اسے زی بن معاومہ کے پان کے جا یکنج فی ٹھب رو رہہ نم دتریکومیرے پا ب لئے ٠‏ 


اہم بآ ےٹوحرتہمعاوینے ان سے یہو اک نے لور کے بیاعضا جو دی ہي 
برہیتی۔ اب یس ان انل کے بد کے پا پھینا اہو کیااس کے لئے بیعطال ے؟ خرتر بی نے فرمایاابیر 
نین اییا :کین اس کے قام لیس عیفر ابا ھی کککتے کے ہوا مھا جا و عب ران مسعد لزا زار یکو لال 91+ ے ول ند مگوں 
نگ کے تھے اس ےحفرت معاویہ نے ف مایا اس لیڈ یکا مر ہیں دیتا ہولح ک ارگ اولا دسفیدرنگ چیدا ہو داقن 


۱ : مور وٰ ہیں اجنیں ول انڈ صلی علیہ یلم نے فرت فا کور دا تھا آ پ نے ا؟ ین الا بر ور کیا راتا کے نام سے 
پ7 زاوکردیا پھر تقر معادیک پا ڑا تے۔ : :۰ ٠‏ 





يَمْناصْلايكُمْ رن تَجْمَمُوْا بین اَخْتيِيِ الا مَاقذ لف ان 
الله کان عَفُوْرَا جیما ۔زالنساء ۲۳)- 
اہ رای نو ںک لیاں زر یکین کش یک رنگرجہوگز اٹ شک لان والا یا ے۔- 





...ایس سے عبت ی لکل مکنا نکی کور وس کے۔ائد اع چان ےاورڑضا گی اعم سید سمش 











فیوضات رضویه (مم) 

ہاور پڑت پر بوتے ؤں می داقل ہیں- ا 

فرما ا کیگو رش تہارے جیا ںکی ج رپ سے ہی ا کامطلب ین ےکیھارے پے وی ہیں 
وٹ ے گنی لے پانک ندہوں جس کو متضی کے ہیں رضائی سے اض ال اور لات قَذسَلقف کایطاب ے لزا 
ایت ہم ا لام سے پیل جوددہو کش کر ےھ دومتاف پ اور تحخُورکُمم فان سے بیمطاب ہے ک وج کم 
ایق کر پا ہواودا نک پرد رش کرتے ہو ولا ان ے مال ہکرتے پواو وا ولا دی اھ ہوا ےان ہیں 
سے ہی 

: رضاگی مال اود ضا شی مم نکی حم تکابیان 

تہ ین ارس راخ یلم43۶ لہ تکالی وت مانكُم المِیْ 

آرضعْتکُم َاَحَوَنْكُميِنْالرّسَعؾعرَيِفَزلم عليه الَْة ولس طَِخرم ین 

7 ضا ما يَخْرمَ مِنْ لاب4 ) × ٰ 
تھا ١‏ 

دی ا۶ یاں :ھ0" رضاگی مجن کے سا تج (شاد یکرنا ائلے ا کی یل اتال یکا ینان 

ہے !وہای ای جنوں نے ہیں دودھ ایا ےاو ہار رضا یی باج ا کی یل خی سم 

فربانگاے: وا ُایسرسول سب لسر زان 

قہاءاضاف کے زد یک مدترضاعت٤انیان‏ 

الا فافل علا مٹیم الین مرا و داد ضکی بریلوئی علیہ الرح کک در ےش خودر یک ف ںیل 
دوزم وھ یا22 پاکی را کے ساتةوحرمت تلق ہونی ہے شی رخوار کی عدت یرت ما یلیڈ شی الزع سز“ سیا 
اورصانین کے نز دیک دوسمال ہیں شی رخوار یک مد ت کے بعددودھ پیاجائے ال ےرت مطلفیئیس ہو اللغ نے رضاعت 
(شیرخاری) کون ب کے قائم مقام کیا ےاوررورھ پلانے وا یکوشیرخوارکی ماد اورال٣‏ ایکوش خوادکی نکر بای طرخ 
دودھ پا کش پرشیرخوارکا اپ اورا یک باپ شی خوارکادادااو را کی بین ا کی ھٹگ اور لککاہ ربچ جودونھ پئی کے سوااور 
اوت ہے لی ہوخوادد ڈگ شیرخواری کے پیا ہداپاائس کے بعد دوسب ای کےسویے بھائی ین ہیں۔ 

اوردددھ پلائ کی ماں شر قوارگی نال وأ کیا بن اس کی لاوس ش برسے می کے جو یئ پیدا ہو دوش رخوار ے 
بای پھائی بن اود کس شوہ رکے علاوہ دوس رےشوہرسے جو ہوں وہ ا کی سوحیلہ بھی بن اس میں اصمل یدیۓ ےل 





7٦ 




















[ فیوضات رضویه (بلم) 





را سے دورشت ترا مہ جاتے ہیں جونب ےرام ہیں اس لئ شی رخوار یراس کے رضا گی ماں باپ اوران کےکی درضائی 
اصول وفرو سب تام طیں۔(خ ان العرنان ,ضا ۳<) 


حمت رضاح تکاعمت نب پ رتا لک نےکایان ۱ 
0) تفر تی ےروایت ہ ےک۔دہنولالڈرسلی ارڈ علیہ دلہ ریلم نے نما کہ انڈتھالی نے جورشتے نب سے رام کے 
ین دہی رشتے رضانحت ہ اترام کی یں ال باب میں حقیت عا این عا ۷م جیب گی ردایت ہے ۔ بیعد یٹک 


نے( جائع تہ ندی: جلداول:حدیٹٹم 1152) 


ٍ۲ 7 ٍ 0 کو و مات ۰ ھ 
)٣(‏ رت عائکشہ سے ردایت ہے کہرسول انڈی٥کی‏ علیہ ول ملمٰنے ف بای اتال نے رضاعت بھی وی رش 


تما کے ہیں جودلادت نت رام سے ہیں۔ بح یٹ نچ ہے مھا ہکرام او مرا لعل مکا ای بل ہے اس مل ہیس علا ءکا : 
اتقاق ہے۔(جائ ترنذی:جلداول:حد مم 1153) 


حر مت رضاعت ۓتحل یہن نی مرا ہ بکامیان ۱ 
رت عا کش سے دوایت ہ ےک بھی رے پا ٹیرے رضاگی چا تش رف لان اوراندرآ ن ےکی احجازت چا کیاءٛش نے تھا 
رسکی الشعلی دآ ٦٤ھ٭ھيي‏ پیل اشطلیدآ لم نےفرمایاد ہار ے اکا 


وائل ہو سے ہی ںکیوکہ وذ مہارے پچ ہیں رٹ عائکشف ماتی ہیں میس نے عون سکیا رسول انڈی٥لی‏ ال علیہ ول زلم ایت 
وق یہ 20 ٠‏ یی 
نعورت نے دودھ پلایا ہے مرذ ےکی لآ پ نے فر ایال چا ےکہوھاارے پا لآ جا ٹیا لیک دجتہادے بٹچائیں سی ٠.‏ 


دیون انف صحابرکراماڈر ریگ فلا کا ا نی ہ ےکر انہوں نے رضائی رشن دانے مرد کے ساتے ہونےکوکر کہا 
بل ٹلم نے ا کی از ت دی یکن پہلاقول ذیاد وت سے ۔(حائع تنری: جلداول :حد میٹ مر 1194) 

رت اب نعبال سے ردامت ‏ ےک ال ےعوا لگ گیا اکیایکیشھ کے پا دولونییں یں ان می سے اک نےلکک 
اوردوم۔ ے نے ایک لڑ کےکودودھ پل کیا ال لڑ کے کے ہنی دولئڑکی ال ہے نت ان حا نے فرماا نکی لکیونکیغی و چیک 


ہی ہے( لین وس دونوں میں کے ساتیحب کرت ہے) یمردکے دود ہکیافیر ہےاس باب می بجی انل ہے امام امداور 


اسحاقیکا نی قول ہے۔(جائح ت نڑی: جلذاول:عدیٹلم: 1155) 
محرزنات رضاح کیأخحجیللکامیان 8 

حرمرت رضاح تالق جن سط رح دودھ پلانے وا گورت ے × ہے اسیط رح اس کے شو ہر ےبھیا ہوتا ہے دودھ 
نے دانے الس کے راگ ماں اپ اورا اع کے اصول وف رو مرام ہیں ۔تواودواصول اورفرو ظا ہوںیارضا گی ہیک دودھ' 


نے وا یکا ہش (شوہر )سے پا سے پچ پیداجو ہا دددھ پلانے سے پل یل کے بعدیادوکوزت کی ادرک ردودھ 











فیوضات رضویه7جلشم) 
پلا ےنسب ا دودھ نے وانے کے بن پھائی ہیں اورا نکی اولا دا کے بھائی پبنو کی اوھ ہے اودردودھ پلائے وای 
عورت کشوہرکاھائی ا کاچ اور کی بن ا کی وی ہے ادرا کا پھائ ا اما موں ہے اور کی بن ا کی خالہ 
ہے ایر داداادرداریاگم ہےاودرشاعت مس ممسا ہر تنگ ٹا بت ہوک یت کردودے پلانے دای کش ہرکی کو دورھ 
پن دالے رام وگ اوردو ھپ دا ےکی بیدا تام ہوگی اوک مال یی سا ۳ ۱۳۳۴ء پوت س) 
ڈو رضاعت می شہار کلت یکم پ8 
تقر ت تن حارث نے لکرتے ہی ںنھہدا کت ہی کٹل نے بعد یٹ خی ےگھ یس نک نکجیرکی ٹج 
وم سن لس میں ہروس ا می ت ےت دلو کودردے ' 
۱ پل ےلین یس نے نیک زم ال علی لہ مکی خدمت یں حاض ہوک لک یکر نے فلا ور سے لاک یا ایک _ 
مادنا اتآ ادنگ مک مس ےت دوفو ںکددودھ لا یا ہے ادردوکھوٹی ہے ۔خق کت ہی ںک ہپ نے جمہ بر چرہ بھیریا 
7 می بجر پل ای لم کےسائناورآ ارت لکیاد :وٹ ےآ پنےفرا جن کزالکا دی نکیا نے 
مم کو صن ۹ 
حد بیثعقیہ لن عارث شیج ہ ےا ادگ یحد یٹ ائن ال ملک سے اورو وق بن ارت ےن کرت ہی اوداسء 
خی ناپ مری کا ذکری لکرتے پل رائس ح یت یس بیالفاطیھ ینڈس ہی ںکیت ا کور ما بھا ہیر رکا ا7ء و 
7 کدضاعت ک وت کے لیے ای ک کور تک کواسیفائی ہے۔ 
این عا ککت ہیں بیس صودت ہی کان ہ ےکا عورت ےکم جا ے ھا ماھداڈانھاقکا می قول ۓے ضس ول 
مم رفرماتے ہی ںک این فور تکگوا یکا نیس جک ہزیاد ہو چاننیں امام شان یکا می قول ے۔ 
پاش جن ای ما دا ڈو کیا ال کہا نکی او یداش ز رن یس ط یف میں ماضیمترر 
کیا تھااین جر مع کت ہی کراب ا ملیکہ ٹےکناکنش نے م کسی لعل +7 ای مغ کی او ںکو پیا ہے این رج 
سے ہی سک نے چاروذ کن معاذ سے سنا ےک و کے فز دی کبھی رضاعحت کے لے ایک موس تک یگوہ کاٹ ہی نین گر 
اگ گورتل اگوی سے اپتی ید لیکویچنؤڑد ےق یکین تق بی ہے۔(جائع تزی: اجلراول: یشنم 1158) 
رت نا ےکا سب رضاعت ور بیبہ ہو نے کامیان ٠‏ ا 
ام ابودائدعلیالرہاپی سنلد کے ساتق رھت ہیں رجحخرت زنب بخت ام مسلمہرشھیالقدع نما سے روایت جےک ام الین 
حنرت ام یپ شی الڈرتہانے نب تضوسلی اولرحلی ول کم سے دریافتکھاک کیا پل ا علی ول ڈی مو ری من نر 
ہے؟آ پ لی زلم نے چا کیو ںات ؟ بیسآ پل اعد کا ےن عکر مھ تن پل 



























فیود / : تشریحات عدايه ( 
اشخلی 1آ لہ؛ کم اعطرتا ہے 4چ اککیائ ال باتک ہن دکروکی دو وش صرف مش یتآ با عی داز 
کش ہول اوریش ا راک کرو کاک یرکیب گان م شال ہوجاے جیرےساتھ خر لآ پل ال 
7 مکی ذوقتش) شر ںآ پ ماع رلک نے راد ہی رے لیے عا لس ویک ( مکی اک ساد وہ 
بنوں ےکا جائزکل ) لی کر) ام یرٹ کماکہجھے لو ہوا ےکآ پملی ال علیہ دک نے زرہ(یاذرہ) بی 
ال مکمھ ےکا کا ینا دیاےآ پٹالشعلید ہکم نے جرت سےدریافتڈرا کیا لرگ بل درد ےامجیر ےکا 

۱ پا ںآ پک اید پل نے فر میا یر اریہ ےادداگردو ری یھی ہوئی ق تھی ددمی سے ددد شیک بھائ کی شی 
ہے دوفو پمودقوں یں وو میرے لعل یی لہذ کسی ا کی جنجرکی ہے دوخلذ ے) مھ او ای کے اپ اس 
ٹڈ نے دہ ددھ پل ا تر رے لے ای ڑیوں اور و نشی م تک رر سن اداد :جاردم: حدیٹن مر 291) 
دو ںوی نک رن ےکم تکایان _ 






پ۹( قرف لو تا ره ان کو یزیالررلزر ار 
اتيف مہو زائٹر) 


٭ نو ںکوئیائ یش یا میک کین میں صحب تکرنے بیس نی کیا اسکتا۔ کی دی اتا ا یف ران ے* ا 
کیم دو و کو کرو“۔ ا سکی دیل یا اکر مکی لعل یفراندے' ”ٹس انال ارآ شرت کے دن پرایمان 

رگتا ہو اچ نوہ وہنوں کے تم مس شع مک رے۔ 

دویچوںکونکائ یش ککرن ےک یمان تکامیان ۱ ۱ 
۱ ان فیروزدٹھی ےک لکرتے ہی کان کے ولد نے نھب اکرش نیالی لعل ول مکی خدمت میس حاضر: 07 

عو کا یا رسول ای ال یدلہ لم می مسلمان وکیا ہوں! رم رے کا می دوش ہی ںآ پ نے فر بایان دوفو شش 

ےن کو کو چا هواپے لپ نح بک را یع یٹ فرب ہے ۔(جا ئن تنگ جلداول:عدیغنر 1134) 

دوہنو ںکوگا جم عکرنۓ کی رم ت پیعلف دطل فکااجما ا 

صا تا ۲ن انم او رساف وخاف کے نا وکرامکاجما حم ےک دوہبنوں ےآ اک ۔ات فا نکر اترام سےاود یڑ مان 
ہواوراس کے یا می ووکیس ہو ں وا سے اققاردیاجاےگاکہ ا کو برک نےاوردوس کو لاق دےد س رت 
پڑےگاجخرت فیزوزفر رات ہی می جب لان ۱م ارام دق کی جا یں می کنی کی ہی ںآ تحضر لی 














فیرضات رضویه (ملٹخ) 
ای علیہ یلم نے جرد کان یش سےای ککوطلاقی دےدو۔(مندا) ١ ٠‏ 

. ماجرابو داد اوت غدکی یل گی بعد یٹ ہے تر خرکی و سی تی ا عی لم نے فرمایاان می نے جنے 
چا ہوا ککورکلوادد ای ککولاقی درے دو اما تر ری ان کت جس ران بیس ای شر اش کابیاداتگگ لکن کت 
شاک بم نف روز یکنیت ابوقراش ہواور یو اتا ایک تی ہواوراس کے خلا ف ہکن ے ۰ 

حفیت یھی نے رسول متقو لپسلتم سے عو کیانکہ بارسول الڈ لی علیہ یلم می ای وی یں؟ پنے ریا 
اع سے جے جا ہو ای ککوطلاق دے دو(این مرو ) یس دی سے مر اکٹ بن فیروز ہیں ریشی اتال عنر یجن کے ان - 
سرداروں یں سے تھے جنہوں نے اسو نشی تو نک لکیا تن ڈیو ںکوجزڑ ہس م گنیس ہوں ایک ادخ أکرناان 
سے و کر اچھی رام ہے ءال کی دیل ای ن7 یت کا وم ہے جو یں اوراوراوڈییں پہشقل ے 

صحفرت این سعودسے ا ںکاسوال ہواةآپ نے گردہتایاساک ین ےکہاق رآ لن کن جو ہآ یت (الا ‏ ساضضکت 
ایسمانکم ) جو :وشن نک ےہار دائیں پا تھا الک ہیں ال پرحضرت این ود نے فرمااتبرااون گی تیر داتئ اھ 
کیککیت میس ہے جو رکا اق ل بھی بی اشمپورے اور ار بعر و بجی بی فر مات ہیں وٹ سلف نے ال مل میس وف ٹر 7 


یت 





جحفررت ان جن مفان سے جب بیستلہ بے چا ایا آپ نےفر مایا ایت اط لک رق ہے دص ری تام میں ڑا 
سے کرنا سای دہال ہے الات راہ نی ایک صلی سے طاقات ہوگی ای نے ان ےکبھی کی سوا لکیاانہوں نے فر مایا لگ رھ 
سپ تی ہوتان می ای اکرنے دان بر تناک ہزاد تاء ۱ 

لت امام مالک فرماتے ہیں می رشان ہےکہیفرمانے دالے خالاع یکا ناماس ل شش کہ بدا مک :لن مروا کا 
مصاحب تھااورانلوگوں پآ پکانام پھاریا پٹ تاتھاجفررت لیا بن عام رکچ و مل نے حعخررتگی بن لطاب ےسوال : 
کیا رمیرییعکیت میس دولونڑ یاں ہیں دووں٦ٴ‏ پس ۲ گنیس ہیں پیک سے میس نے تاقات ا مک کے ہیں اودھیرے ہا 
الس سے اولا بی ہوئی تج اب مرا چاہتا ہ ےکا کی بن سے جومی رک لونک ہے اپ ات قائ مک و تفر ما ہے ش یت 
کال می کیا ہے؟ 1پ نےفریا یلو یکو اوک کے مرا کی بن سے مینعلقات قائ مک کے ہوہ ای تن کاو رات 
کے می ںکہی ا سکا نا کر ادوں را کی کن ےل سکیا ہوں ؛ ٦‏ 

تفر تہ کم اہ ججہ نے فربابایکھواسفصورت می پھی :رای ہے دد کہاگ را کا اود ات طلاقی دےدے پااتقا یکر 
جاے قد راو کرت ارک طر فآ جام ۓگ :ےآ زاوکردہیے یس جی اتی ہے ء پگ رآ پ نے می را با پککرفر ما یتو زاو 
عورتوں!پدلونڈیوں کے ا نیا حلت وقزصت ک اط ےکسا ہیں ہاں الہ تد اش فذرقی ہےىشنآ ذاوورٹس چارے ز بادوقع 
کت اوراونڈ یں می سکوئی تعدادکی قیرکیس اوردددھ پل ئی کے رشن ےگبھی اس رش کی اد دق ممکو رج عرام ہو ال ہیں جذْسل 


۔ے6*لًََخک٠٠‎ 


















فیوضات رضویه (ملاتم) 
اور بکیاوج سے تام ہیں- 
یا می مات تع ےت لا عدوخویر 
توقف اول الکلامعلی آخرہ فلا جرم یقتر نان زنورالاہیاں ۔ 8 
کلام کا ااو لص خرکی یرم وقوف ہوتاےلہز اروف جھےاول وآخرزرانے میں مقترن ہو یئ 
الکانوتہے۔ ۰ ۴ 
ولا یجمع بین الا خین ۔رالنسای 
گی نس کے ول نے د گی چو ںکواس کے ایاج میں تع روا پڑھا ای ہنا نے وانے ت ےکا“ 
اجزت کاخ ہذہ و ہذہ ' برانے اس اوراس کے یا کی اجازت دئی۔تدوٰوں ےنتا باٹل ہو جا ےگا کیو کی 
بن کےا کا اجرارکلام کے خرکی حصہپرموقو ف تاور خری حص یس ا لک ذدسرکی ئک نکا کا کا اتاد ہے چک دو ہو ںکو_ 
نام کر نام ہدایز باہش شی بچوں سے اقرارکاح کیو سے دوفو ےکا ہائل ‏ کیا ۔ مکی ہین ے 
گا کے ال ہونے گی وہ یہ کہا لکا لگا کلام ک ےآ خرکی حصہ بر م قوف توااو ری ےکا قرارشرما اٹل تھا ومن ٠‏ 
١‏ ملقوف علیہ ہن کی وے پاٹ موگیا ۔اوردوس ریا نکا ما گال رونا ےکر ےکیے ا رس اقر روا طرح 
آ خابتکرا شاباش تا ہزادرفوں ک1 پل ہوگیا۔اود یا عد ہگ نابت ہوگیا_(ردں 
.وو ونیفرکی با نکی شاد انم 
۰ (قوز نَرژعِ مُت آکول گا روي می یکغ4 لِصدْرو من اَغدهِمُمَ٥ارٹی‏ 
مَحِلہ ط( و٤‏ اِذَا جار طلابَک الم وَإِنْ کا لَمْبَا لْمنكَوَْحَةٌ 9و المَنگوُعَة 
َزطرءهُعُکم ‏ لی لْكُزْعَاَينع الا رك عَرَم رز 7 
انب یذلا لعنكُزعََعكم الع , وکا المكْوْعَة گن زط 
الْمَنلزْكة یقدم الع وَطَكَ ِ لَرَفوَقَة لِم مَوطُوٰءَه مکحم و 
تم و 
27 روٹس نی ایی ٹون ےس اھ شا یکر نے جس کے۔ اتد دو کرت ا یا درست ہوا کے 
الما ےئل سے صادرہواہےاورا کی ہمت ال کے لکی ط رذ رف ہاور جب پردرست ہوجا ۓگا پچ رو ہنس ا سکیٹ ے 
اتکی ٹن کز ےگا اکر چا نے انی مکلوم کے ات وی نکی ہ کیو کو یور گی ا ار ے موطو ‏ ؛ کشا ہوگی _ 





تشریحات عدايه 


2 





ہے و سڈ ھ ے و 








فیوضات رضویۂ ( (یلاٹم) 
ےت ٹس کو سے ایی وٹ کر ےا 7ے کنا لاذ مآ ےگ'الب تد اگرووموظو :( ّ_ گر 
ےا ا م کر ایس کی ویر ےو صوزت موہ ہکوہ کے تو لکرسکنا ہے کوکشم بی کے اقترا رے 
جع کیصورت معدں ہوجا ۓگ  .‏ ٹس !بی لوج کے ات کر از ہے اگ راس نے ( یلو ( نی بکے ات یکم 

کیو اس صورت می بھی وٹ کات ہونامعدوم ہے کوک رق ق (لم یکر سی یں موی 
دو انی ںکوش رن کی مت اع امت ےت 

حضرت قبیصہ ین ذ ے ے سسفرت ھا 
درست ہے ایس ضر رت عتان نشی ال عن نے فا اکا گآ بی تگی رد درمت ہے اوردو گآ تگیردبے درستش 
نمی ا سکو نی کر روٹس چلاگیااورایک اورشھالی تٌ ملاان ےآ بجی مستلہ لپ چاانہوں ےکھااگریش خاکم بنا 
یکرت تخت زایا شا کاٹ ککتاہوں دہحال ہرک زوا ےگا الا 


َ روا ت نہ 


حضرت امام ما لک نے فرایا:! را نے ایا :دہ انکر ےکر کان ما ' 
یسمش ےجب گ٤‏ گزگ ناقاخ ط(الگؤ سیا ظام ےیاکدے۔ 1 


6ہر۔ 


.لصو طاامام ماک :جلراول:حدی نٹب 1009) 
شا یں دوبان بیو ںکوش کر ن کی عمائعتکامان _ ٠‏ 

تی شی اعد ےگا وت مس تی و 
آ نے فر مایا ارڑیں/ھآ یں میںئنیس ہیں ایک عی وقت ش کر کے ان سے ماش تک ربا یک آ یت ےترام ہوتاہے اور 


دوسرکی سے علال ححضرت ای ن۶ا اس فر مات ہیں لو یں جھ پرھیرئی راہ تک وج سے جوان سے سے نس اورلونڈ یو ںکوترامکر : 


تی ہیںفیکن ای خو رآ یں یں جوقرابت ہوال سے بج پبترا کل ہوٹ٘یس ؛ جاہا لیت دا لی ا نورق ںکوترا مم جن ہیں تر 
عم جح ہراپ با پکی دیو یکوجوا نکی گی مال ضہہوادردد یو ںکو ایک سات ایک وقت میں ٹیا یں کر و وترا کی کھت 
تین اسلام نے7 ران دوفو ںکواگی تما قرارد ای وج سےالن دفو ںکاحومت کے ہیان کے اتد فر مادیاک فا0 
ےو ہو یرت این سعودشی التواگی عدڈرباتے ہی ںک ھا راو رتس تام ہیں ددی ڈیا ںچگ تر ام ہیں پا ںقراارش 
میکس ن1 زوین چارےزیاد وشن کر مت لونڈییں کے نے بیعڈل٠‏ 


حفر یھی بھی بی فرماتے ہیں ا ریغرباقے میںحرتثان اتی عدنے ا بارے مس جو مایا دی لف ٠‏ 


گی ایک اعت ئگ یکس ہے جن میں سے رت این حا گی یئن ادا ت2 ا ںکیائکل یس خودا کی حفرات سے بب ت سن 


کک کے لی 
























زیوضاترضوبه (۸) ...ری ...تق بٹب 
لف ہواہےدعسرے پک ائ و لک طر فجحدار ناکرا نے مطلتاٹہیں فر کی اور داےقو لیا ال ٹ٣‏ 
پ ضرق وفزب تا منتبا ءا کی سکخلاف یں موائے انچ رجنہوںنے الف کے سد ارگ دخ کے اغران 
ےم حدکی اخقیارٰے۔ : ٠‏ م یں وت ٦‏ .1 
اورالاجما کی خالف تکی ہے کال لعکم والوں اور یج بے والوں ک2 انفاقی ےگ دہ بی ںکوش رع ما می جن 
ہی ںکر سک دواوٹ یو ںکڑھی جآ یں می ںی ہوں بی لیت کیایں۔ ینا می نویس لا نے ای طرح سلانو ںکااقا 
ےا سآ یت یل ماس می من وہ زا می ان ےم طرح یا رام ہے اور اکر ڈیا منکر تم ۱ 


ہوں ز پھ یجلسی اتا طٰترام فرش مکاح اورککیت کے بحدری دونوں عالتوں شل ن یسب کی سب برا ہیں ء ضرا ت ٹا نعگ/ 


کیل جول علال تہککییت کے بح یل جو گل علالِ ایر یک بی کم ہ ےک دویہنوں کے عکرنے ساس ادردوضرے فاون 
سے اہی کورت کیاکی ہوا کے پارے میں خودان کے جو رکا بھی بی رہب ہے او می یل ان چنرجزانن ری ضنداورز 
کال جت ےالفن دوبہنو ںکوآیک وقت نا میں رکا بھی مرا اوردو یتو ںکولطوراویڑ کی پیک ران تن مناجلتا بھی رام ہے۔ 

ایک عقرمی دد:ہوں سے کا کا . : ۱ 





7 


طقن تَروَج تن فی مفتْن ولایڈزی تھا اُولی فرق زی 
ضَة اتا اط بیقیںہ و وَمة ری الین دم از وی اید تَعالَجومل.' 






َ‫ ر گھ رو ہہ کے دو اھ ور نییں سر اک ا 

و فععَْنَ الفرِیق طوَلهْمَا ِصْف المَهر4 لنه وَجْبَ للاولی . 
منهْتَا, وَنْعَدتث الَزرِكهّلِلعَھل بات فْضْرث الَهمَا ء رَقیِ للا بد يِنْ فی 
ُل وَاحِدوِيِنهُم لھا الڈولی از الا يِجَمَال لْمنتَِقو . 


تر 


ارکو ٹن ددعقروں یں دوبہنوں کے سان شاد یکر لا اوراسے ہہ پیل چا ان مس نین کے سماضھ 2 
شاری+رل ے تو اس مرداوران دوفو ل نوا ان کےدرمیا نگ ند اکروادی جا ۓگ ینان دونوں مل ےکی یک کاأاں 
زی طور بر بامل ہے اٹ نک یکوئی صورت یل ہے کیہ پیلے ہون کا یی چلنا رنہ یی ای ککونا ذزآرارد ہی ےکیکوی 


صورت ہے یوک ( پل )ہل ناسک وی ف کر ےکاشموناے پا یوضر یدگ لین ہو چا ےکور : 


ان دونوں خواقی نکونصف مب ر ےگا کیہ ران دوفْول مل سےکہکی والی کے لے واجنب وکیا تھا ورس کے پیل ہونے سے 
ل بی 1 وج ےپ ہونے ےک سردم ہکان صورت دونو ںکیطرف با بے گ ئ : 
یکول کے مطابق روز ہوگا ان دوفوں می پرایک ہٹوک ےگ رای کے ساتھ نا ہواہے با راس بات پہ 











اتقاق ہو جائۓ' کیونکہال خ کاپینیں ے۔ 
ذو نو ںکوڑکا ہیں یش کر نے سےتحلق فی مال : 
ایر نے دوپویں سے الیک می عقد یس لکا کات کا با ال ہوگااوران دوخو لکوان کےشو ہرسے جداکرادیا جاۓ 
گا اور رب چدائی اگ دخول شق جماغ سے پ ہوگ یت ان دوفو ںکوہر لود یں ووایا جا ےگا اوراگر دای دخول کے پھر 
27 زرل اود لین یس سے ج سک مقدارکم ہوک دوان دینوں شر سے رای ککودیاجائیگا۔اگ ری نی نے دوٹینوں سے 
خنلف ریش نشی ہے بعددیکرے میا حکیات جا بعد ہوگادوفا سد ہو جانا اورشوہ کے لج ضرورکی ہوگاکہ داش ے 
یں رگ اخارکرےاگر ددخود ےماعدگی الا ردکرےاور5ا ای یکوا س کا ال ہوجائۓ زا ای مور کرارے۔ او پھر یتو دگی اگر 
دخول جا سے پیل دا ہو مدکی کے ایام (متنمبردعدت دغیرہ) یش ےکوئ یحم نازڈنیس بداو گر دخول کے بعر 
مدکی وا ہوقی و مر رنلمااد دہ نین جس سے جس کی مقدارگ ہوکی دو نل جافۓےگااور+ می پرعدت داججب ہوا راگ بے پیرا : 
بہواف ا لکا مسب شابت ہوگا- ۳ 
۱ راخ کواتی وی یی کی کور نے اس وق تب ک ماع ورہناہوگا جب ک ککہائ کیب نکی عدت پودگی نہد جاۓے 
اوراگ ین نے دوبہتوں ے دونتٹروں یس یی ہے بعد دتکرے نیا حکرلیانگر مو می ںکیکس بن سے پی اورک س بن 
سے بعد نیا عکیا نیودت ماشو رکم دیاجاےگاکسددیا نکرےاگرودیا نکور ےک فلاں مین سے پیل او رفا ان ج 
بن سے دی ناج کیا تھا اس مان کے مطا ٠‏ لکیاجاۓ (ی یب ۷ا کا بای اود در یکا نا باضل قراردیاجاے اور ٠‏ 
اگرشو ری مان کر گت بورقضی ان ددفوں جی ےش ہرک مع درگ کرادے مع دی کے بعدان دوفو ںکوتصفمہر ےگا بش شی 
دوفو لکا بر۰ برابرہواورعقد کے وت ضلین وواہواور ینید ھی بمااے وا 2 بوئی ہواو اگ وو کا ررابرن ہوان ' 
نی سے ہرایگ گودوسرے کے ہ رکا عقال حصہ ےکا اد راگ رظ کے وقت م تن نہ ہوا آ دھھے مب رکی بجائے ایک جوڑا را 
دوفو ںیا جایگا۔اوراگر یدک جماع کے بعدہوک تب را کو کام را ا : ' 
اود پمف ہنددالیفریاتے ہی ںکرمتلہ کور ہکا مال دقت واج ب کان ددوں مل سے پرایک یو یکر ےکہ بی 
جھ سے کا ہوا تھا ارگوا وگ ایک کےچھی پا ض ہوںق دوفو ںکوصف مبردلایا جاے گال ن اگ دووں بی ںک نیس پکرمعلوم 
وی سکرام می ےس کا کا پیل ہوا پاذان کے پارے می کول یمان سکیا جا ےگاج بک ککسددو کی ایک بات بتلن 
77 کرٹ اود دنو کے یاصورت یگ کر وو ددفوں قا کے پا جاک یگ فک ہپ دوفو ںکامرمارے اون 
داپ ہےادر ار ےا مطالہ کوک تیسراولوی داش ری یں ہے( من ہار ے خاونذ کی ود ل وجب ہے اس میں ہم 
دووں کے علاوواوڑی تس ری حور تککاکوئ یق یں ے) لزا ہم دووںل٦‏ الباتپماقاق/ نل ہی ںکشفپر۔ نے فیس اس 
کے بعد قاضی فیملِکر ےگا اوران ددنوں مم تے چرایک نے انا کا پیل نے پرکواوڈیٹی سے مردیرتصف ہب رواب 


چا 7ک 








فیوضات رضویه (ملنم) 


پیا دلو ن کے درا کردا جائ ےگا کم تام لا کا نفاقی ہے نیز دو ہیں کےےسلسلرہش جوا ام بیان سے گے میں 
دو ای تھا مموقول شی بھی جارکی ہوں گے ج نکا شاک ایج کوک دنت اپنے ا میں رکنا) ترام ہےاوداگر یھ تی 
نے دوہنوں سے ایک قد یس نیا جح اکر اتاد یئا ہاشگل ہون ےکاوجہ سے ان دوٹوں بنوں اوراس کے درمیا نگجدگی 
کرادئیگی لنادوفول بنوں کےمعدہہوجانے کے بعدیجگران دوڈوں جس ےس ایک ے با کناچا نا ںکرکا 7 
رٹل ماناے پک ہوئی ہواوداگ جرگ جماع کے بعد ہوک یا زس صورت می دونوں بنو کی عدتگزر جانے 
سے پیا ںکرن جا نیل ہوگااوراگ راک عرت ش ہےاوددوس کک عدت پور ہوگئی اس بن سے کا ِکرت چا ہوگا 
جوعدت ٹیل ہے دوس ری سےا تک نا 2 رنج نوس ہو گاج کک امن 71 عدت لئ نبا جائے جوعدرت ٹل ے 
ساوداگ رک سے پان ول شن ےم ایک کے سماتھ جا ہریت وا ئن سیا کر جانا ہوگاننس سے اع 
و کا تااداگرا لین ے ملا کر ا ےش ے جما یل ہواھا) اس سےا وقت کک ہکا عکرن اننس +وگاجب 
تک ای ما نکی عدت پوری ہو چا ےکی نے ما ہوا تھا ہا کرای نکیا عرت لپرگی ہو جائۓ شس سے جمارح ہوا تو 
ران دوفو یش سے جس سے چاسے نا حکرکناے۔ : کے 


ا دای انی ں ئک اش لآر ہیں سے ٠‏ 


شس ضر بیک وقت دو :نو ںکواپے نال رکنا جائزنل ہے ایر بیک وقت دہ پاندی بہویں ےئنس لیف 


اص لکر ایی مساس دہ حکرابھی انوس ہے( یی ریش کی کیت یٰ بک وقت د اود کی ہو دوان ٠‏ 


دوفوں ذذ حاصلل نکر ے بگران مل ےکی ایگ جیاسے مساسی و جھا وخ رہکرے ) کیوک ران ددقوں مم ےکی 
ایک ےی للف لی کے بودووسرکی بن تام ہو چا ےگ کی دوسری ین سے ابی وقٹیأی لف اس لکرسکا ہے ج بک 
کی بہ نکوا بے ا خر مکر نے۔ ای راگ اٹل نے ایک باندی خر یئ اودالی سے جما حکرلاچ ضس کے بعد ا کن 
کوخر یدک تصرف بکی ی سے جا ناکرا ہے ددم کے جماح اس وق کک تر ام ہوگا ج بک کفک ہبہ یکواپے لے ترام نکر 
نےاورتراممگرنے دکیصورت ہل ہےکہبا ےا لکااں کرد بااپتیککیت سے کال دے با اڈ زاوکردے با یگوہ 
کردے پافروخنتکردے یاصدقکردے اوریامكکا تپ تادے۔ و 

اس طمرش ہے بات وط فی اہ کریفس حح کو زاوک کل ح کو زاوکر نے کے متراوف ہے( مکی نے ابی 
با کی ےکک می نے تا 1 داحصہ یاتراچوٹھائی تص ہآ زاوکیاق یگ لکوآزادکرنے کے مراوف ہوگااددال سے جما کہا 
ااوگ) ہیطع اس کےلتن ححکو اتی یت ےلاک لکوا نی کلیت سے ڑکا لے کے مرادف وگ ۔اکرصرف بک : 
جا ۓےک ہیی بج پرترام تا ںکوکہرد نے کی وج سے دوسریاے جھا حکرناجائزکیں ہوگا جیا ارک کےپیش وا ٦ارادل‏ 
روز وکی یز سے دوس کی علالپں ہ جال ینیج سر گر ایک مو تض وخی کی حالت مد ترام ہو انی ان ا لک وج 





ا نج 














فیورضات رضویه (طمثم) _ 
سےا لک دوس رق بن الس ہو جائی اط رح فا 6 ا حم ات 7ں 
کاانیں‌ے) یں 07 : 
دویو لکونکاب مغ اکر ےک مائدت نی جات 
7 اکر یئ نے ان ددنؤں بہوں ے جا را جوجود ہا نک ا ںکی لیت یقاس کے بعدان دوڈوں شی ےن 
کین اتھ خأننئن کرکنا ا شیک نود بلاطر ین کے مطابی دوس یکو اپنے ل ےترام ضنکر نے۔ 
یش نے ان دوفوں پا خی یں یس س ےک جو بیک دقت ا نکی لیت می تھی سی ای ککوفروشتکر دیا الین دو یی 
حی بک وج ےلوٹ/آ گن ا کو ہبرگرد اتا یکن اپے جییکٹخ مک کے اسے دالیں نےلیا یا کا ا حکردیاٹھ انگ زی کے وہر 
نے ا نکوطلاقی دیدگی اور کی عد بھی پور ہو ان وقوں یش دش ان جس ےی ایک ےجھی جمائندکرے " 
ایک د سی می نکواپنے ل ےرام تکرلے۔ 
میٹ نے ایک باندی سے کا حککرلیا وا کےس ات 2 8992ء2039م+( مب نکر لا اس کے للخ وی 
ہوئی نی ےئ طف حا لک رن جائزٹیس ہو اکیوک فرش ]شی زوش کا۱ جیٹس فا سے حابت ہو جات ہے لے گر 
و گی ہوئی انی سے ما کر کات اج ےگا اکا نے فرش ششنی ز وجب تکاا شخحقاقی) مم دو یہو ںکوّ کیااورے 
ہے ا 
رین نے اپب نک ے جا غکراددا کے بدا کا بین سے اح و ہوگا اور جب نکاح اہو 
گیا تاب دہ باندی ہے جما نکر ےگا از چرابھ یت کمکوعرے جماع کیا ہواورالمنکود سے ال وتتکک ما]دکرے 
ج بک کک ابی ا ری حکو مکی کو کور بلط ریقوں یں ہ ےسیا ایک رید ے اپ ل۶7 ام شکر نے او راگ راس نے 
انی اد کی جن سے اکیاصورت می ناج ا ہاو کے یں وا یا نگ نے ارگ ے۔ 
اش نے تی با نوا جا کے بعذا کی بن سے یا عکیلر دو یا ںی وع سے فا صدہوگیان وج مکاح سے 
وو ند ترام نہہوگی ان فراع گے بعد ہنگوحرے جا عکر لے بن کے جھا کر ناعرام ہو جاڑگا۔ 
اکردوبچوں نے می سے کہا ہم نے ازع ر ےگ ھمارےساتھ لا ہیا حکیاادد پانفاادوفو لک زبان ے 
: ایک ساتھدادا ہو اور امیس نے ان می سے ای ککا جیا قبو لکرل ات یا جائے ہو جائگااوداگہ پیل خو دا نس نے ان 
دوٹوں نوں سے کیا اکن زم میس خ راج ایک کےساتحد اک برا ارہ پک ےو اتا نا حکیا اوران شی ہے ایک نے قول 
یک کر وف ںکا امراف ہوا 
اما حرف رات ہیک تر نے انا پیا حکروانے کے لئ ایک1 دن یکواپناوکیل بایادذر پچ کی دبصرے؟ ر٢‏ گی ا یکام 
کے ے اپنا یل ار لوان دو مر سے ری ےا یرت ا فا ان عورت ںکی ٠‏ 
٢...‏ ل7ل کم 

















۷: پچ 
ضات رط 7 
فیر ات رضویه (جرتم) 


: کر ےکیلاقی کے ووسرے ون میرم شک کے اعضاءپوزے تھے اط ہیا 


اجات کن نیرگ رد دبع مل یمعلوم ہو اہ ووونو ںکورٹس رشا ٠‏ یس میں نین وس ں5 نان عثا 


الا ایک ماتھاداہوۓ تھی صودت مل دوفو ںپورتوں کےا ہوں ےی ش رئاہ دو ں نیا ئ انگود ںآ 
اچازت ےہول یا اکا جات ےاورائی کی یراز ے47 بی کہ موگا۔ ٰ 

شا زونے و و او انل ےیک مک نید 
شوہ کےطلاتی دی 
ہھگا۔ 


بب کی وی ےاگی دت دن ارز تی الیظور 





7- ۶ 7 : 0 : 
زی میانے ای و وضو زمر ٹم ایک طلاقی ان ان لاق سی دی یا ناذا ہو جان کاو سے نا 7 
کے یائارت ست چنا کرلیافرضیکہان می ےکس ای صورت کے پا ہو کیج ےد ورشکرندت کن 


دی ہوق یس کڈ ات ای کی بین سے دہش ای کاو رس کی کا ماج تن می ا نکی 





ہے ٹا کر اوہ ایر اکا ی١‏ ناشلا نے ےا راج لے ادہش ٠‏ 


سے باددد فو ک نیک تی ایک کے اھدنا ام و (عااس کےزادعدت ما ںای سے ناکرا پائ 
21 ۷( اور ۱ 


نکی کک زان تی ا کے علاد وید نپ روس ےکا کرای حا گی _ : 
,"0090 نب۰ ا کی رت پورگ کو جائے الک 
بن سے شاد کر نا چان زی لوگ الہتاام ا ولیفہ کےنزو دای نزاوت مال کا۲ رارق ےنا کا 
چان ہوگا گاج بکررسا ینز رت لام و وف اورتقرتٰ!یا مث وج من ب 
ےکی میا نکرسکماے۔ 
لد کت مرش مق لکاتار ٰ 
ار یٰشو ہر ک۰ا کی می رگ مہ کے کیا کی عدرت سز ہدے ہو لڈام ہک کر انان 


گگیاہیں) ا رت می دھا جا گار لئے ہد ےکا رم ہوا ے؟ ام ا فلا دن ہو ےکھوڑ ارم دا . 


خی م عرت اہی ہے او کان کی قش راقو سس ہا رح کی مغ یو ل۷ ارات 
لپن ہیی سےقائل اقبارن: بگ گر سد اکر ےم مر مت پل لہ کال ہے یا 






لا یراتا رکز رکا ہو ورای یل عدت کی ہونےکااءکان ہوا ارت اپ 
یسام وجود 0 شک تقو لمج رہوگ اورا کی لے یک ذقت ارد کوک سے پا سا وگ 


پان 20۷ 
7 نعل فو کت میں ا سس 















نو کا ببدی مر ہوکردارافھرب بی جا جنوش ہر کے لے ا کی عدت وی ہونے سے چلال یا ببکن سے نیا 
کرن ا ےیک راس کم جا ےکیاصورت ‏ ا کان سے ا کرناچائۂ ہے پھرگر دم رر وودتمسلیان ہوگردار 
ارب سے لوٹ اورائ کاو ہرائ کی بن ے تا کر چا انگ نکا ما فا نیش ہوگا اور اگردہ ین کے سساتح اح 
ہونے سے پیلد ٹے تحت انام ابویفہ کے ند یک تو ا بصورت بھی ونس ا کی ببن سے نیا ںکرسکتا ےلان 
ان شی ضر ت امام اولیسف اورضرت اب گمیفر بات ہیکرش ای صورت یش اا کی ہن سےا می لکریتا۔ 

٦‏ اگردوبینوں ےقاودوطاحد نیا جکیا تق دوس ری کا نا فاسد ہے اورا پر ارت لام نےءاو رارقا یکو موم وہ 
دوفو بیس کر یکروے)! رود ؟ یکووخولی ےق لگقر: وکردیات میا ککاکوئی 07 بت ہوگاء 

اوراگمرائ ںکودخول کے بحدجداکیا را کو پرد یا ہوگامشل او مقر وے جک ہودوواجب بوگا اود پعدرت وگ اور 
نب فابت ہو گا ءاورکہلی سےا وقت تک مج رگ اختیا کے جبکت دوسریی کہ نکی عدت شگزرجاۓے حا نی شش 
نے .۔(ناز ی ہد کاب الا ) 
عورت اور کی مال یھی ھا ٹین یکوفکاح می بت کر ن ےکا 

رلیْجَمَ بب المَراؤ رَعَعهَا از خَالیقَ از 

اکا رتا طلائُنگخ المَرة علی عَ لی خَاليقَا ولاعلی ابا 

َلَعَلی ابد أَخْيهَا " رَهذا مَشْھُززء تَغْززْالريَدة لی الاب پیل : 





مہ 
خی یج سسمنھھفسف تک ۔امںکی 


وثل فی کیل ال علیہ فان ے: ے :کسی غورتں کے ساتداورا کیا پچلوییا کے ساتھ یا ا کی خلل کے رات ا گا 
بھائھی کے س ات یا ا سک یی کے اھ (بیک وقت ) فا ندکیا جائے راچود ادا لوکیت گی روایت کے 
ذد یناب( کیم براضافہجانڑے۔ 


مم 
00 تن و ا لہ یلم نے فرب ا یاعورنت کا 20 بھی پ 


اور نگ یکا ای رجا ابی طر سی گور تکا نا اگ خالہببادرخالکا میا ای بھا گیب نکیا جاۓ اورتہ بڑے 
ا کے و یکا نیا عو رنے نا چرولی انہک نے ا حدوال یکا نیا بڑےناحددالی کیا جاۓ- 
. اض زس نا ودا ور ہر حد یر 300 مریث77) 











فیوضاأت رضویه (ملرتم) 
)0 تصںظسب جس ات ل ےا یرود 
ای ا ناکرنے ےا فیاہے۔(سض وو :لم :حدمفٹم 301 مریث217صمدم(ی]) 
8 ( )رت ا میا تیاغ سے ردایت ہ ےک رسول یسل لعل :1 زلم نے فر یا یی ادرطا کت کرنے 
: ےاوردمالا نول کے ککرنے سے اوردوبچھوچھیدں کے مر نے سے۔ 
سن ابو داود:جلردوم دیشر 302 حدیث71۶ حدمدمآ) 
ین ام رآ ین تح قاع دوخیر یق" 
طرل‌يْجمَع ب ین امْرَآتیي و کاٹ اِخحداهُما رَجُلا لم بَجُز لہ ان یزوج بالآخری) 
لن الْْجَمْع بَْتُمَِقْضِی انی اطع وَالَْرَابَة الْمْکَرِمَةُ الیگاج مُعَرِتَةلِلَْظع ء لو 
ٰ گا الْمَحرَیْيَةَُيتَهمَ يِحَبّبٍ الوَضَاع يَحْرُملِمَ رَوَیْتَا بقل ۔ 
تمہ ا 
(ؤائ‌ش ۷ ادگ کا نیب مکنا اگکران دوفوں میں سےکوئی ایک مرک روح وی ہل ن ہوا 
. کردوددرکی کے ساتدشا دک لے۔اا کی وی یے: ان دفو ںکوڈا مج کر ن ےکی صورت می ر جت داری کےتقو قکی 
االلائمآ ک ےگا جوقرابت کا حکوما قراردچ سے و ملع گی کی تا قر ربق ہے اگ راع دونول کے ورمیان 
حمت رضاع تک یرے ہو گا دا گا کل دا ےپ کچ یں۔ 


مس ت لگا کے عارشی ذرا لع واسباب: ٠‏ 
الگح: 
8 یجمع بین الا ختین ۔زالنداء ۱ ۰ 
انام دو ڑوں تی اکر نام 1م بے صاحب ہرانک ارے میل اعد وککعت ہن 
٣ ۱‏ ...2 
لمع پی امراء نین لو کافت احدو لا لالہ زا دہ وین ع٢‏ م ص 
سر دھلی) 5 
٢‏ ید ودنا کن شکاجاے اکران من ےآ ای ککوم سو رک ہیں تھا لکا نا دوس رک کے سا جائز ہف _ 
۴سدخول پھاکی بی اما نکوش عکرن: 


سےے۔__ 











مك ئ اتاءکغ التی نہک ۔(2كا:۲۳) ان بیو یں ے جن سم مع تکر چم 
ا یک پا نکی پھویھی یا خالکش کرنا: 


خخرت جا بر ب نکبدائف نگ شی اوتع کت ہی ںکرسول القد ہی ںو فیس اتی دک با کیپ بھی بادگی 





ے.۔( صن نی ٠‏ ۲ ول 1۸۱کت ارہ قیتان) 





چا کہ نے : " لا 
مسلمان مرد کور تےکا یا کافر ہشٹرک رہ ور سے چا اف رمرددقورت الا کو لک یت اح 


۵_لعررازداخ: 

٠‏ ش کی چاد ہیدان ہوں تو ا نکی انی لکہبارتوبل کے ہوتے ہون ےکی اودورت سے کا مر ےکیونکہ لام 
مل چارگورناں سے بیک وقت نیا کی اجازت ےیلیک ناکرا سک یکو وی فوت جو جاے یا نے یکوطلاقی د ے دی وو ١‏ 
از عرت نا حعکرمکنا ہے فور تک یم ہےک ویک وقف من صرف ایک دی ا برق ہے ا موم ہوتے 
نوتے پآعدت داکی ہدتے جو ےکی دوس ےمد ےکا ں کی اجازت رکیل 
٦٦عرت:‏ 


: رو طس می سیت : 
2 6اک شیا عورت می کی اوزم رو تع نے مگ ری عرت ری ہو جا ےتوب رفکا حکرنا عطال ہوگا۔ 


ںیہں وت 
وحلائل.آبناء کم الذین من اصلا یکم زالنساء) اور تمھّارے نسلی بیٹوں کی 
پیویاں رتم پر حرام ھیں ٠)‏ ۱ سن 


نم۸ .نی رککتی می مرمت: ٰ 
سی سک مار چ چا - پک مغ اکنا 
۹-رین: 
جیورت ےا عکرمیاا ور وکا ےا کر اع ہج۔ ٠‏ 















5 نات رضویه (جلم) 


:غیرد خول۔کا ما ےناب 


کا ہنی شا ما نکرتے یکرت زیدبع ایت شی دش ےسا لماک این نے ایک 
مرن ےگا اید الاک ال جانے سے پا داکرد یل( فا مکردبا)کیا یش مکی ا ںی ماں ےڈا ) 
ڈول یی حضرت بین خابت دشار عنہنے نر مایا یں ۔( مو ایام ارک کا طوصلج نار یّہتان) 
|١‏ رمفقوداشو ہرگارت سے ناج : : : 


سعی کن صےاب بیا نکر تے ہیں تعفر م گر بنا طاب شی اش دعشرنے خر مایا : مس گورتکا اون لا پبت ہو جا اود 
اس کیمعلوم نہک دہکہاں پارسال۱ کے اما عد کزارے۔ یروہال ہد ہا ےگ ۔( سام 
ال ل٣۳۳گھجاردیہتان)‏ 


۳ ۔ لا خلا شردالیگورت سے ناج : 
نے او توق دک اوس مد کے بھی دای ںکرکا کا اد تکاطال× 


ہاے۔ 
خفرت ز ہیر نع بد اشن رشی الشعنہ میا نکرتے ی ںکصول ال 090 پلایل 
تیمہ بت وھ ب کون طلا یں دیچیں می ال کورت نے عبدانشن جن زہیرے کا کیا نے بدا رشن جن ز ہہرنے ا کورت ٠‏ 
۱ سے اع راف کیا کیوک دہ سے چون ےکی طاقت ئل رھت تھے یی انہویں نے اسے اک رداق رفا عرنے ال یگورت سے ا کا 
راد وکیا کہ ال فورت کے پیش ہ رت پچلرانہوں نے یی متلہ ول اد لک سے دک رکیاتز آپ نے ای اورت ئا تا 
کیالودفمایا:دوتہارے لے علا لیت یکہدو لی دوسرے سے 0 الک میس ۳۰۵ مت فاروت 
ثان) 
۱ 00 کے اصول فو ضا ہیں: 
یور تکڑگہوت کے سات رس سکیا ہواورو وش کی اش رگا ہو کے داخل حص ہووت سے 7 00 
تما وجائمیں گے ۔( درختار ءال ۱۸۸ء1 ا رٹی) شا بہاں پرقرمت سے مراامرمت دای ے_ ۱ 
اعد ادا نگ یتقو : : 
.نیش ود تکواپفٹس علوفاو ما فکاران کے توق داجہاداشبہول گے اے اج 
نئاو اگرکر گی یسور تکرامحٹ بک ہگی۔ 


لے 








7 رضویه(2 بمخم) 
۔کر رخف مرجشن سے تو زکر کے لی نک با جب نو اے ٹیا عرامملی نی سو 
فاوجرے ات 
۵ا جو نکی د۶ یشادی: 
ع۴ ےشوانم کے نز دک نو نکی دوسری شادی چا نز ں کیک ا یک ون بھی ضرورت کےعحت میا ہو ذقی 
لہزاجھ چزضردرت کت مرا ہو دیدرت ای موی (۷ا۷2) 
٦‏ بینتقید ولوگوں کے ہا اح : 
دواک جنہوں نتم وت کےمقیر ےکاا نک رکیادہ ہا رے لک می مرذزائی یا قاد یا اسوسس ھت 
مل اورشان رساات ملل یذ و نآم رکا می ںککنے وانے دو دن بندکی +د پل لی ءابلن حدبیث ال اش اورا نکیا اتا غکرنے 
ون ےلوگوں کے پا ملرانو ںکوشادی ہیا ہکرت ہرز چائ نیل _ 
ہواریی حالنت ہہ ہوجگی ہ ےک لوگ دن کے مواطلات میں پالکگل ہی دل: 20‪ 
رید گے ہیں کہاگ ری ناب کی شاو یکرنی ہو فی جب براددگ سے با ہیں رش کر ہو تی کی جاتی سے 
کرل کے والو کی قومءان کے رح و روج ن جن کے رٹ انز ان کاو بای حالت وکریہتفذاومگھ یلو اف را دی 
تا وراش چائیبا ٹیم بش اوراس کے بحدشکا نام رک شرائ ادخ ری اہن یاں اور مرائل ت ےکرنے کے بعدیی 
لوگ اعتا کرت ہیں پچی یبن لوک پک یھی ادتما کی لکرتے کیو ہایک ہک یکا ند یکا منلر لین صداغسوں :یلوگ اپ 
دی رماویٹواہیاتے وقت پاب سے دی نکیاعلیم حاص لکر تے ہیں اس کے بارے اتتاپھیہ یس رک ےکیراس کے ان مم کر 
کیابین مگمرا و ذرقوں کے عق راگ رلوگو ںکوسعلوم ہو کی اودانصساف کے ساتھھ لو کتھفی رک یی ق یرد نیاد لو بن یت :وہابیت اور 
اب سے پاک ہو جاۓ سیاددہ ےک مک شر فکآ خرکی حد یٹ مارک ہے کحفرت این رب نافرماتے خی کہ بعد یٹ _ 
تم دیکھک کس سے دبین حاص لکررہے ہو لق نی مع ۲ای ۹۸۹ ءکتہفاردقختان) 
ریت رضاعت کےسب بی کامیان 
فرلابَاس با مجْمّع بَْنَ امراؤ نت تع ام لا ین ل4 نَا قرَبَة عق 
َلَرَضَاع .َال کر بَا ور ابْتة الژز ج کو تھا دكَرَالا َبُوْز لہ الَرَزْء 
بامْرَأق بی کلت :فركا اپ لز رز اکر جن رخ یٹ رط ا 


سے کے 


ُصَوَرذِلِكَ من کُلِ جَابِ 











مہ 


ُ اس کو ابع یں ے ارت اوداسی کے ساپ یھ ہرک مو( جشھ ہرک دوسریی ود سے ہکا می 0 را 


جا ےکینالنادڈول کے درمیان کو ترارتٰڈ باورضاعتگرأشن ے۔ 
امامزفرینرماتے میں :ایل ہے کیونہٹ ہرک ہکا وپ 1ر ا 2 


ساتھشاد کن جائکل ہوگا۔ ہم بیکچے ہیں :ا پک بیو یکواگ ر7 پکگ ا کان کے لود ت کہا ظا ٦‏ 


چائا ہوگاادرش رط بی ےے یورت دفو جا مد پا ال چاہ۔ 
: شر : ا 
اضطل بے بلہفاب ش ہر بی دڈنودو ںکاشخ کر ناترام ہے' وجن یس سے ہر ای ککوم رن لکرنے سے دس رک ای کے لج 
عایض ہو یی ےک پچھویھی + ای گر پھو یچ کومروفن کیا نپا ےن چیا ہوا ای اس پرعرام ہے اورا ری یکوم وف کیا جانۓے نامرا 
یھی اس پرترام مت دوفو رف ے رارف ے وق شا تام وگ می ےرت ت ورای کے شوہ رکڑگ ان 
دوپوں کشخ کنا عطالی س ےکیونکنشھ رکیل یکوم روف کیا جا ےتذاس کے لئے ا پک کا جرامرۃقی ہے مگھرددسری طرف 
سے با کی تن شو ہرک لی یکواگرمرد فی لکیاجاۓتوریاشمی عوگ٦ااورککی‏ رشحدعی ضر ےگا۔ 
۱ رب کینشردطخرصتکایان 
زی یدگ کے پیل نماوند ےل ۔ ای حیمت شردط ہے ۔یشنی ا سک ماں ےا ماش تکر لمات رہ سے 
می ےااحع تا ماصورت دگرعلال رگا ۔فسی جو رکم(دہورہیہ جن ہار کرد پروش پائیں ) بیقیدااباوال کے 
اقبار سے ہے بیورشرطے کی ہے اک کسی اوریھی زم پر دش یامخم ہوگی تب بھی ا سے ٹکار عرام ہوگا۔علال يہ ٠‏ 
علیل یئ ہے برحل یحل(7٢)‏ سے نعل دن کس فاھلہے۔ وھداس لے کیا ےکر کال (جاے 
ام) نان کے توق ہناش جال خادات یا رتا یگاد رام لج 
کی عورت اورال عورت کے پیل شوہ کی دوسرکی یی سے ہونے وا واج میں کرنا انز ہے کیکلہ 
یہاں اک وت اود نکی کے رمیا قربت یارشاعت کےاقبارےکوم یس ہے 7 
ہا امام زفرکی دا لف ہے: ان کےنززک ا اکر ایس جے کیک یفودت کے پھلشو ہرگ دس رکاىوٹ 
: یب رگا کہا ےس کے لے رت ماقوڈ/اجافشجل ىیگیاف ک گا گا 
ے2 زاس صورت می ل1 کاب نکرد:ضائیلڈٹ جا:اجد ۱ 
اس کے جواب می نف ئ٤‏ جات ان ا2 جارخا ہل انید اسول یچ یڈ 





س 





لہ تج 
أرفیوضات رضویه ممامغ) (ہ“4 





فرن کر ےکی ضصورت می شائن دوفو کا ٹیس شی ںیک دوسرے کے ات ماع درست نہد ہا سور رہ یہال 
اگرلکیکو رکذ کرلا جا نواس کے لے با پک مکو کے ایا عکرنا درس تل لی ناگ رپ یہی پہ 
اکور تکوہ کر لیت اتب کا رٹ کی بٹی سے ا وڈ یں ہے ادا ور تک رف کے 
کیصورت میس ا للڑکی کے سات میا مکرن جائز ہوگا جی ضا یکا تقاضاىہ ہے :یعدم جواز دوفو لططرفے پایاجانا 
7 ےا لے ڈرکورہبالاصورت بیس شادی یکنا اوران ددخو ای نک کر ناجمارے نزو ریک جانڑے۔ 

ناک ذر چم بے مھا ہر تکا وت 


َال فَتَيْ رَنٰی ار حَرُمّث عليه اھ وَنّھا 4 ررش و :انال وجب 
خْزمَة ٤‏ الْمْصَامَرَةِ زی یَعْمَةفلنتَلَ بِالْمَحْظُور 


رَََ اق هَُطَء سب جرد روا ا ریت یی کل يك کٹل 
تََصیْ ولف وَفُروْعُیَ َاْصُوْلِم وَفْرُوْعه رَكَذلِكَ لی العَکُس ء کیٹ 
بالمُزو عَرَملا رصع شور هی العْطوۃ٠‏ .وه عمق عِث اه 


صع فآ" 


سَبَبُ اون لا ِن عَيْکٗ إلَه تا 
تمہ ۱ ۰ ٠‏ 7 
جو کسیاکورت کے اتھ نا وکر لےقذ اور تک ماں اورا کی نی لس مردپہترام ہو ای کی ۔ امام ش انف راتے 
ہیں :زناء کے ذدر یچترصت مصاہرت ٹاہ تل ہو لی کیونکہ رای نمت ےنس لمنویکام کے ذر نیت ھاص فیس ہوگیا۔ 
ہناگی یہ ہے :و کنا" جم“ ہونےےکاسبب بےاولا دکے واسلے کے ات یہا ںک فک ہا لکانسہد تک جاۓے 
گی ان ددٰوں میس سے ہرای کی طرفٗ مل طود پت عورت کے اصول اورف رو اس مرد کے اصول اورفرو عکی طرح 
ہویں گے ای ط رع اس کے پرغلاف ہوگا اور جز' ےحمل لکرنا حرام ہے ماسوائۓ ای اصورت کے جب ضرورت 
. لا ہھ۔اوزددموطلوءہ ہے ڑی قرم تکوخاب تکرلی ہے ا اخقبار کرد وا ولا وکا سبب ہے ش کہا اغقبار ےک ہو ڑنا 


ہئے۔ 
3 


حم تمصاہرت کا متخ ںکایان 


رت ای نع ال کے مہ ںکہاز رو ے ضپ سرات رتو کی عو یں مرا مکی میں ۔ اوداز ہے منما ہرس بھی 
ات شتو لکیپجوزٹ تا مک گئی ہیں پچ رتعضریت ان عبا نے یا مترحَمٹ عَلیکكُم ھنم 4 ۔اشار: 











[فیوضات رضویه (طلۂم) تشریحات عدايه ٢‏ 
3) نرک پڑگا۔(بفاری)(سعگووشریف :جلرسن: حدیٹٹر .392) ۱ 
ازرو ےنب جوسات رشتوال یکو رٹ سترا را ای یگئی ہیں وہ یی ماکیء شا ءین ؛ گی مخال تنگ بھاتی۔ 

مصاہر تک آتریف یکا یان ۱ ۱ 

مصاہرت ال رشن اورقر اب تک کچ ہیں ج ماع کے ذ ری ہائم ہو اور سے سسرالی رش دگھ یکہا جانا ہے چنامچہ 
مصاہرتىإنی س رای رش ری وج سے جوسات گور ترام تر ارد گی یں ان ش سے چا رق پیش کے لے حرام ہولی یں 
سکہالن سے ےک ایا حا می اوس یی وقت ہا ںکرنا جا ئ ریس ہوتااوردہ ہیں وٹ کیا مال مشقاساسلء بے اور پوتے 
کی بیو یاں نی ببداود بت بب اکر چ دو کت دی یچ دو ہکی ہوں یسے پڑپوتے اور وتے وظیرہکی بیدیالءباپ اور 
راواکی بیدیاں اکر چادیہ کور ہک ہوں جیسے پڈداوااو رکز داداوی رہکی بی یاں ءاپی اس بیو کی جن جس سے جم گر 
کا ہومسزالی رشدکی وو جن جو رٹ جو ہمیشہ کے لے مر انیل ہیں دوریہہیں ہو کی جن : یک بچھویچھیء بیو کی خالہ- 

ححفرت ان ع با نے اپتی با کی دیل کےطود رق رآ نک رم مکا 1یت ھا چنا نا لآ یت می نی رشتہوال ان 
ساقوںگوزت لک ذکر ہے چوترا قر ارد یں اورسسرالی رشدکی و سے جوگو رت رام ہیں ان یش سے اک کا ذکراس 
آ یت شس ہے رکآ متاوں ےرخزمٹ عَلَيْكُم نم)4 ۔اناء29) 
کا بت کے ذر بے ما ںکی حرمت میں فقہ ش انیل یکابیان 

ما یی عالرحم انی ند کےساتی دک ہیں حعخرتممرد بن شیب اپ ولدادردوان کے داد تیأخ لکرتے 
ہی ںک نب یک رب لی ال علیہ لہ یلم نے ف ایاج دٹی سیائورت سے یا حکرے اس بح تب اکر ےا کے نیہ ای 


عور تک کی ے کا کر جا نی ںین اگریحبت نہک ق ا ورت می ا کی بیس کے لکیےعلائل ہے اوراگرکولی ھ 


شض ا افورت ےا کر ےت ا کی ماں اس پترام ہوالی ہے نواو ای نے محب تک ہو یا نکی ہو لام7 ری فراے 
ہی ںکہائ سی حدریٹ کیا تدع یس ءا نامیعہ شی ؛ن صباخب اوردہٴ مورک ن شجیب سے دواجی تکرۓے ہیں اورای نلمیتا ار 
وونوں حدبیٹ یں ضیف ہیں ۔ اکشر بل مم کا اسیا حدیٹ بین ہے دوفر مات ہیں کہاگ رکوکی نک شمیعورت سے میا 
کرکےاس ےےبحبت سے اخرطلاقی دے دےتذ ا لک اس کے یی علالی ہکان بیو کیا ماس ال سور ت شش 
ترام ہے چا ہے دوال کے سا صحب تک کے طلا ق رےپااس سے پا لک دلل الا ارشادے وَأمَّاث يَسَايکُمْ 
(تجہ) اویہاری دیو ںکی ما مہارے یرام میں امام شانتی اج اوراسحاق ہکابھی می قول ہے۔ 

: ُ (جائ تر ذریءن اءث افریثٹ١۷۷۸)‏ 





[ فیو ضات رضویه (بلاٹم) 
زا سےترعم تما ہرت کےگھوت لہ نی کے دایل ا 

امامامذرضا بر یلک فی علی ال رح ہککصت ہیں را مکی یھر کوک پا امیاں ان گور لک بیاں جن 2ئ 
نےححب تک پچ گر نے ان ےحبت دک ہق رونا پئیں۔ 

ا ںآ برک مشش زان مدخول۔کی امام اتی اود مض طرر ذف "لی فی حجور کم "ما 7 پل 
پاما ماش رطع ت مال ۔ ما زیو یں سال والیعورت سے نیا حر ےاوراس کے پیل شور سے ال کا ایک ا 
پایسلہ تح کے -پھگ اگ یسل گا جلٰرکاولے ٠‏ 
بھی نا حکرنے اور مادر خر دونو ںک تصرف شل لااۓ- 

لاالہ الال یر پرکزشر/ یتر رسولاڈیسلی ارھالی علی: یر یں ای مر یف نسائکم نان خلا تکا 
زوجہ کون مہو نا بھی پالا تھا اق شر نیس کیاکی لی ماں جٹی دوٰدن جن سکاکنیرشری ہوں اسے علالی ہے بردوفوں نے 
تفع سس علیہ یلم ےکس دج لیر ے۔ 
عالائکہ پرکزکنی ری "نسائکم ' میں داف یش را نکی میں پہ 'زبائیکم "'صادق: غالبا ان ترامو ںکوعلال بتاۓے 
ہویے رمقلدسا ح بھی شرن رک ری ا جابت ہوا ثحاح جع رح مسق آ یت "فان لمتکونوا دخلئم بھن" 
تحریم نٹ کے ل یکا نی ٹیس :نی ش رط وض ردریچھیانی سمینی نہووعلتہ ہے تہبتزوعلت ا بآ بوکر یں ند ہاگ *النی 
دخلصم بسن امش ان ئود نز کی بیٹیاں جن کے اقم نے عحب تکی ہمعلوم واصرف اس فند رعلر تک یی ہے اور یتما 
مرضی یٹ ھی اب تکہدد ایل گورت ہے شس کے سادا نے عحب تک لمکم71 یت ا لک یٹ اس پترام موکئی ڈیر 
ا کی ای با رات یش ےتولیزشادے۔ 'وحلائل انسائکم السذین من اصلایکام رام گنی تپ 
تچھارےائن بیو کی جود میں جیکھا ری پشتدے ہیں- 

کش یر "الین مسن اصلادکم شی یکا ںکی پشت سے ہناخ ران اص فک لین کافاع 
یرہ دنہ کے واسلے لونی وصف "ال یی ٹ ےکی جوروہونابھ یحو ظذ یں ےک یردخ لی شردرترام ہے اوردہ 
اف لی مش دائ فئس ءاوراگ راتا امن می ج ے پعلال اذا ب مد ریم در اکپ ےلت تام 
نیس جن بکک مدخول تو می عال"”وامھات نسائکم ' کا ےکیترا ممیت ھا یوق ںکی ا جیں۔ 

یاں ھی وصف زوجحیت قی نی ںک کی مدخول ہک ماں بھی ہیل پور بالاقاق ۱۶ع بیع ای رٹل 
ے"ولاتدکحوا مانکح ابا ؤکم من النساء ''(اباپ ںکطلدووؤں‌ےفاںاد/ہت) 

بس اگ رثا یی عق بیجن عق خی رقیراوریکنی وٹی می دہ جاراشان جب باھ لہا سب واشع می نل نظ ر 


آر ہس ئتت ئ یں ےی ےہ ہہ ۲ 


٦ 


















لو پر و 7 
فیوضات رضویه (طلرمم) ۱ (4 تشریحات عدايه 5 


صرف دنولہ ہوا اگ چا گانارں,اپ"دخلمم بھن موب عز دی نے دخول علائل وا مککوئی ق رزگرد 
فربای اور اں ے١‏ طلاق ٹیش دوڈوں داشل ,تو جھھدی بیس ہورٹیل بے کرےاودد لی لکہاں پگ ول۱ ال کےخلاف 4 
اکم کیا نے اپ دص تصرف حال تج یا ناس یاصوم مااکاف باا تام رنحب تکیہ کب ال بنا 
امھ رام نہکوٹ عالنکہ یتو تراما بگ ہلا ۓےکرامنے بہت دوصو رت ذکرف ربا می جن مس دشول و ٹول بکورت 
وا کے لیا ئا کیک اوراس سے وی پا تق موج یر خر موط ٤‏ ہومائی ہے ملا ای ککنیردوموی یں 
مرک ان سے جال سے مقار ب کر ےگافش رکیٹراس پرتام ہو جا ےگاء لی اپ لہ کیٹا کی 
کافر وی رکناہ یا پک ا لگورت ےعیامخت جس س ےہا ریا او رفا ہدیا یسب بالا تھا لن دق لک تا تکترام 
ا کرو لی ہے الاک کرات سرے سے خودحی علالل یں _ ۱ ۱ 


اقِل ان مال سے رن مظاہرو امقناد بل تقاتیکا جیا جکنی سک زاس پرخودق رآ ننقیم دییل شانی :ارس < 
تق رآ نم یل فیا کش تو زان مظا رباشبہ نسائکم "یی رائلءاوریحدوگ"دخلعم بن "بھی حاصل بت تطعاال 
گی وش کی مرمتہ شا ہزیر نے ہد سے نیاں کیا تھی ت نما کرک یا ممشغو لپسا ہوااورکفارہتہدیاکیاال : 


صورت ٹل اسے دواہ ےک ہن ہکی بئی بھی اح اکر نےء : 
حاشیفلر یش ری ت مر رسول اد٥‏ اتی عی کو ابع ھاکورتپ ق رن اس پترام ہو اور 
ج بت کفکفارہنددے اے ات لگا نا انز تھا ءلمابت ہواکہ نا شرط ننلکاءجطال :الام متا امت 
صرف وی ہے اورھا ص٥‏ لآ ی تکرب یوکہجم ورت ےےقم نے بیع را محب تک اکم چہبلا ا اگ چہبروجقرام ا کا 
اق را ہگ ٠""۰"ئ۰)'‏ 
زناےخرممت نا شی مہب ارت نان ٰ ۱ 
کی ہمارے ان گرا مکا نرہب+اود یی اکا رما پرکرامہش١ل‏ حفرت امیر الج نع رفاررق وتفرات لا حاہرگرام 
عخپراوڈ بن مسحود وظرت الم الق رآ ئن بدا بن ال وتخرت اق وہای بی نکعب ونخر ت ران ب ن ھن 
وفحضرت چابز رھ برارڈر وتظرت مفت چا رخلاطتعصد یقہ بت الصدب موب رب الا انل الٹ رت علی ہم این 


ھا یئ ازج جات منسن بعر ل اتابین سیر نسیب ویام !برای دم عام ھی لام 


طاوی داام عطا بن یبا ما واا مین ین ییار وا اداوراکا تل امام دا کرای داماد 
یل ا ان بن را ہیاک رایت شی ایام ماک نا کا سے نت نما مین 


: ( وی روب ااءکتاب النکائ ءرضافاونڈششن لا ہور) : 











فیں ضات رضویه (مخم) 
زناسے پیراہونےل کی حرمت م نشی نراہب ارلعہ 
زنس وی بیدا ہو گیا زان رترام ےکک یی یٹی سے اود ڈیا تزام یں می موب الوطیہ 7 
اک اودادب نی لک ہےء امام شالڑی سے وو کا اباحت مج بھی ٹکیا سےا ل ےکرش را ہی ٹیس تی 
کرودرے کےجالے سے پٹ کےگم سے خارؾ ہےاورد رڈ پالی ای را لآ یت ترمت می ل بھی دو دا لال 
ہے الم( ہب دی ےجس پرمہورہیں۔ ا : 
. زنا ےترم تمھماہرت خابت نون میس ائ لفواہرکا رہب 
حاففصلا الد نکھت ہیں زنا ےحرستخابت ہوگی پایں؟ اس میں ا لعل مکا اختلاف ہے ۔اکشر ا یل مکاقول 
ہےک راک یھ نکی عورت سے بدکار کو ال بدکار کی وج سے دوکورت اس پرترام نہہوگی ای ط راگ راپ 
بیڑئ کی ماں(مص) سے یا ا لک جن سے(جودوسرے خاونرے ہو) زناکر ےگا تا کی کی اس پہترامئیں ہوگی 
(دلائل کے لیے د یھت نے لقدیے) احناف اور د نل علا کی راۓ یز نا اکاری گیا عم تخابت ہوجا ۓگ ۱ 
ا شوکالی اورصا حب فقالند نے مورک را ےکوی قراردیا ہے کیو یق ہکآن می ش ای کت بیکھاگیا لماک 
دیو ںکی مان ترام ہیں اورانسان جن عورت سے بدکار یکرت ہاو دوا لک بیوکی نیل بن اتی ہ ےکا کی مال رے 
بای یٹی سے کا تام ہوجائۓے۔ 
حرمات کے کر کے بح دک اکا ےہ واحل لکم ما وراء ذلکم ان کےعلاد وس گو رت شتہارے لال 
ہیں ۔ت رآان کے ا موم نے عبات کےعلادوسب سے کا کو اق ارد یاہے اورلر نے ز اکسا بت می می شا ات 
کیا۔ایط رب حد بی شی لچھی ا لکابیا نکنل ہے۔عدیث‌لایحرم الحرام الحلال ۔ 
( بن ین ماجہ کاب الا ) 
۶م طدلیکیا نکر مد ے <٢‏ بے بیروایت اگر مرا ضیف بے ایل یعرفاے ٠‏ 
جداراستدرلا یئل نایا جا تا تام ڈکودودا لک تام اٹ کیا اکنا ے پانول ج برا کب اک 
اٹرححضرت ان ناس رش اما ےئ ند کےا تحعغابت ہے ان وط السحرام لا حر ادا الیل 
7 زبس ےمم ت اتگل ہوئی - 
ٰ خول زوم وعدم لیصورت یں مرعمت ساس .یل اہب ار لج 
نحفرت ان ع با فرماتے ہی ںکہ ج بکوگ یفص ابی بیو یکودخول سے پل طلاقی دے دے یادوکورت م رجاےتز 











فیوضات رضویه (جلنم) 





ا کی ماں اس پرطا لیس چو“ ےن کے ا ور را چر ا 
رر *عطا ہن بج ول ءا سی رین :اد اور ہرک ےبھی ای طرح مروکی ہے چپاروں اماموں سا تفہ اد مور 
علا سلف وغل فکا ایب ے۔ 
امام اہین جرف مات می لفھی کول تھی جع ا تکا ہے جوسا کرو صورں م رام لات ہیں اس لے“ کہ 
اتکی نے ان کاحیمت کے ناتھوغو لک شریس پا ےکرلکیکی ا کے لے یش اتی ہے برا پاعا 


ہے جھالکادیگی ج ےکسا کا خلا فک رای دقت جا ئل ج بکر چانقاق ہوارای فرب عدیث م لگای 


مردئی ہےگوا سک سن کلام ہ ےک رسلا علیہ یلم نے فر مایا کوئی مر یاعورت سے کا کر ےگ رای نے 
اک مال سے نا کیا ہب ہے سے پل ہی ارسےطلاقی دے دکی ہا اگ رجا ہے ا کی لی نے کا ںکرسکس ا ےہکو . 


۱ ای دی ث کس دکزور نی سنہ کا جوا یگاکت پایا ا ٹس کے اسم ریا اگوا یک 


ضرورت' جگیں_ 
شحبوت سے تچھونےۓے جا ھت 





ج4 َال الكَافِبی رَحتۂ الله با 
تخخ: رعلی کت لوا کٹا ئرا یز رارق رو رکزھارن کر 
. عَنْ فَهُوَو لے َو الْسَیٌ وَالْكر لیم فِیٰ مَتی المُوْلِ نت 
الشُرْم وَالإخْرامْ وَوُجُوْب الاغْيِسَالِ فَلايَْعَقان یہ . 

رلت اق ذمقٌ کرت 6 پای از ھی تزیے اغوں .ل 
شيتَریوا تی رازہ ینوخ وخ وانھڑ کی 






وو گر وم ھر 


× زجب اڈ الخ اکن جيَلنة بالانژال 
یج لح مض لی الین : َعالی ھذا ان الْمَزاَِفی اللمِ ۔ 
ترجہ 


رٹ کرو یحور شوت کے ات چو کےقر اس مردکے لے کور تکی ماں اوخ یرام ہو جائی گی خی ام شا 
ران یں :ای ہو گا۔ سای الا فک یمک گے“ جب دو اد ت وت کے مات ھچ نے ارہ 











[ فی رضات رضویه (مرم) 
تب عورت مرد کی شرمگا ہی طرفہوت کے ات بے سا ام شا نکی لی می ہے ونایار کنا یدونول دخول کے یا سا یں ایا۔ 
کی وج ے لن دوفو ںکاٌجہ ے روز پااترام کے فاصدہون ےےل کے واج ہوئے"" ک ام بت ایس ہوتا تو دوفو ںی 
اس کے اتی تملقی یں ہوں گے 
مارک دحل ہے ہے: جو اود دنا بب ہے ج وٹ یک نے جا تا ہے ۱قاط کے ٹپ نظ ریہ کا قئم مق شمارہوگا۔ پھر 
وت کے سات ون کا مطلب مہ ہے: لہ( تال ) متضشرہوجائے با اظنظار جس اضافذہو جائے ادد میا را درست 
ہے اور اورپ یں امش رگا رٹ ھےک یرف بات ادرف ہی دز ہک جب دو کنا 
کر یہو ہو۔ 
اگکرمردے روا اوراسے اخزال ‏ گیا ایک قول کے مطابن می با تقر تکوواج بک د ہچ ہے تا ؟ -- 7 
الکوداج یگ ش/ِنّ یراس کےافزال کے ذر یئ مہ بات داع ہوئی ےک کل کک لے چانے والئشس ہے۔اورای 
اصو لک ہذیاد حور ت کی شرمکا وی شمحب تکرنے اعم شال ہے- 
حممت مصاہرت کے ذرالج واسبا بکابیان ۱ ٰ 
لاظام الد نی کی ہیں ۔اک رن یک نے ایک گوارت سے جا عکیا جن کا وج ےا لگورنت کے پیٹاب اودہا ءا کا 
مقام ایک وکیا تا کور کی ماں ما کر یوالے کے لے خر امنیس ہو کوک ا صورت می لن کے ساتمڈی سکہا جا سا 
کرای نے عورت کے باب کے مقام ھی یس جما کی ہے ال گر ما کے بعددہوکورت مالمہہو جائۓ اور معلو تھی ہو 
جال ۓےکہ یل نین کے نفد تر پیا تو صورت ا گی مل ای کے ےرا ہو جا ےگ ۔اودینس رای 
حرضت ہما ککرنے سے عابت ہولی سے ای رح شہوت کے ساتحھ ‏ عور تکوچلونے پوسنہ لے اونکہوت کے منات ور کی 
شرمگا وک طرف د یھن سے خابت ہو چان ہے۔اود ہہ ذکودہ زی شی چون وی رد ٹوو فیا کیاصورت می ٹ1 میں با جوا 
مگیب تکی صورت می اورخواہ ٹورک یصورت یس تفہ کے نز دریک بیتیوں جکماں یںمجر تی۶ ونے بی اککھا کا اآلپارے 
می شبراورغیرشہہ براب ہیں اورااس سلسلہمی ںشہوت کےس ات مہاشرت (مردذورنتکاشہوت کے مات الیک دوسرے نے لپن ) 
ھی و ےگ مس ہےامی رع معازہابھی مہ یم ہے ی ےکی رد تک ساتوداتون ےا کا ھی میم ےکشن 
انتا سودقوں یش قرم تا بتابوجائی ے۔ 
ای نےیشجوت کے۔اتومرد کی ذپقص کی طرف و ریبادت کے ساتھاسکو پاتھ الو لیا اس صورت مل 
کی کے اتحوومت مسا ہرت ٹابت ہو جا ےگا او باقی دوسرےے تام اعضا مکی طرف د یھن ہے اوزا نکو کو اتد لاٹ سےقرمرت 
مصاہرت اب تی ہو ہا اگ بد کنیا تج لگ ناشودیت کے ساتح ہو راغ رکا اتلاف کےحومت خابت ہو چا گی 
قرمت کے سلسل ہش کور تک شرا: کے اہی دی ےکا پاش ہے پکگیئمد کے وڈ یھن تےحرمت ثابت ہوارن 























5 نوہ ۲ : - 17 
[ فیوضات رضویه (ملاۂم) یھ تشریعاث مدايه ے] 


چنا یلان ےگھا پک اگریر کک ہو فور کش رک کو دس نواس صورٹ میس تخت مصاہرت فا تل ہو 
گیکیون ارت جم بکھیی ہوک ہوق اس اش کا٤‏ کے انددولی حصہ پنھرٹس پاقی رما کاندرد حص راس وتتنظر 
پڑ کیا جب دہشت ےچک یگاۓے ہو نے شی ہو اگیم رون گور تک شرریاو کےاندرو ح وا سط رح د ھا اکردریان 
م بادیک پرددیاشیش وا ال ناندرولی حر ظرآ را 2 ھی مت بت ہو جن ےگا۔ ہاں اکرش آ یدید ھا 
ودای ش اکور ت یش ظ1 ار نے ا لکوت کے امھ ھا ا مرد رن ال گور تک ما ل۱7 ام ہو اور 
یترام ہوک کیا کی نے شرمگا کی دیکھا گا اکا بیس دبکھا۔اگرکوک عورت پل کے تی ک ےکنار ےپ یا شی ہد 
وی اردنے ا کاکس پالم دیھا چرس کے بعدووشوت کے ساتھ پان جیما کی شرگاءاٗس دیکا اتال 
صورت مم لگگی مت اتیل وگ ال کرادت ایس بواورمردکی کہا لک شرا یہ بڑھ جائے ارات شہوت سے 
اتد یقرت ثابت ہو جا ۓگ 
یس سے ہرم ت مصاہر ت ٹا بت ہو ےکیتھی جئیات : 





می اکور تک شہبت کے مات ھونے سے عرمت مات ہونے کے سال میس بیض رورکی یں نے کرتصدا جھدۓ یی ۔ 


قومتہثابت ہوک بک چا تھا تھے با چا یبھو لکرچھدے چا ے میا کے زبرز قکرنے سے باخوڈی سے چو اوز 
چا نین دکاعا ات بیو بصورت مم قرامت ٹابت بو جا ۓگ ۔ چا گی مردنے جا کر نے کے لئ اپکی بیو یکو 
“ ند ےا اناج )نٹ سےا کا ولک ہکا اور ہوک کن مرکا دا ہت کے ساتھا کی چنیب رٹ اوردہ 
ڑگ بھی جانا ی'قائ لود تی اس صورت بی اس ھردکے لے کی مال شف ا کی ہیوک ہمیشہ کے ےترام ہوجاۓے 
1 7 3 2 : 7 
ای مردنے وت کے اتکور ت کے ان بالو کو اھ گیا جوم رس لے ہوئے ہیں تو تر ت خابت ہو جا ےکی اوراگر 
ہو پالوںکو اھ گا حرمت اہنس ہ گرا لی نے ا تخل کےافی رما بالوں ک ےو غرم تکاہا وٹ اکم 
ہے اک عر اگ رمردنے مور ت کے اش نکشووت کے سا تمخ پ| لا یا قہمت ٹابت بوجا ےگیا۔ ۱ 
برجم قااگیا ےک در تشھد ت کے ا اتحھ کچ اور ھا اقم ت کاب تکردیتا او بارے بل یی با تہگنار کہ 
عور تکاچھوۓے اور ٦‏ اتد لان ے ایصورت لمزم ت میا ہرت خابت ول سے تب کردوڈول کے:ریا نپڑا مال ہوواوز 
اگ رپا اگل ہوقدداس قد باریک ہوکچھونے وال کا ات بد نکی ترارتٹسؤ یٹ ہوئی ت2 حرمت ٹا ب تی ہوک خوا وا سکی 
ہے مردکیشض وتصویل مس ایتاگی یکیوں نہ ہوجائۓ ءای راک ری مردنے عورت کے موزہ کے ہن ےکا جات 


...قرع تاب ہو جا ےگا اکر موزے پر پاچ اہدا یش لکیجرس ےگادت کے پا لک ایی کچھونے وا ےس بہت 





مک سا سو سا لا 0اش و ہت 








[ فیوضات رضریه (ہلث) ب4۸ 
حرص تما بت فوگیے 

کن کوک کا ات کان تا نپا ال ہو مت خابت ہو جا ےگ بش طگ بی 
لوان ہگورت کےرامؤں ایا منڈل کی ٹھنڈرکگول ہو 

ترمت بت ہونے کے لیے شرورپ کیچچونے کے بعد دنک چچتائیارہے چنا چعلاء ھا ےکیاگ ری نے 
شہوت کے ساتحاپنی ہی لمیارف تح بھا اشن دہ ات ہید کی ہا اپ کی ناک پر پڑ گیا اوراس کے اتد غیت 
زیادہ ہی الک یک ماں ین بیو اس مرد کے ل ےترام ہوجا ےگ اگ ای نے انا توف ای بٹالیاو- 

مصتخابت ہونے کے لج یقرط جےک رن کور تکو ‏ تھدلایا جا با لوس لیا جا اوروہ ای لپشووت بواودقق کی ا پہ 
ہے کیک سم ےکمفوسا لکیلڑکی اب شوت ہوقی ہے ا ےکس ۲ناخ کسی مردنے سی ایک نبال کی سے جھا کیاجوقاٴل 
شہوت تہ ہو مت حم ت خاب ت نیش ہوگی 1 اس کے برخلاک اگ رقورت ات بوڑ یا ہوجائۓے کال ہدوت رد ہا دوخرمتخا ہت 
ون ےکاباعت مین جال یٰ س ےک یوک دوممت کیم مس دائل ہو پت اور اپ ےکی وج سے ال کم سے بارس کت ج بک 
نا الاک مرمت ک ےمم می داخل ہیی ہوئی- ١‏ 

جس ط رح مرمتعابت ہونے کے نے کور تک قائ لشوت ہو رط ہے انی ط رع دکا ای تا شووت ہوا شرڑے۔ ۱ 
رارسا کے پان مفل اپے با پک یو اچ سو تی ماں سے دا عکر لات ا کا وع ےترم مسا رت خابت 
یں ہوگی لیک ناگر جا حکرنیوالا ایا بے ہویجشس کے؟ مر ھا ود جا کر کت ہز نون سکاوج یحم ہوگا جباغ کا ہوتا 
ہےاوراس پارے میں علاء لھا ےکہامیے نچک پان یی ےکمدہ جما کر نے ڑا در وجو رت ں رف ا کا میلان ظاہرہوتا 
ہواورگورٹں اس سے شرم مک ری ہوں۔ 

مرو پالا جو ںی چھونے اور یک کے بارے می پوت می چیا نکا ہو رط ہے نین کور تک اھ لگانے پوس لیے 
ایشا کےاندرولی ح کی طرف د کے وفت اگ شہوت ہوجب حمت نا بت کیہ ااگر دولال چرس ا شہوت کے اتی 
جامیں اور یعدم سخشہوت پداہونو عرمت خاب ت نیل ہوگی اوشجو تکا معیارمرد کے لج می ےک اس کےحض ہن میں 
اییتادگی ہ۲جاۓ اوداگرالیتادگی پل تی ت2 اس می زیادتی ہوجاے ۔اس مہرم مج قو لی ےاودای نی ےاہذاگر 
کسی مرد کےک فیس میں این تار می می حالت ممش ال نے ای ید کو اپتے پاش لی او ب4 رای درا ن یر ا سکاعضو 
خصویش ا سکیل یکی دونوں راتوں کے ورمیان واخل ہ گیا فو اس صورت مل ١‏ انان کے فص کی ادستادگی میں زیادلی در 
پا ہوئی ہوقھ ال لٹ یکی ماں شی ا سکی یئ اس کے لن مر امیس ہوگی .اد یہو تکا معیادال مرد کے لے ہے جو جوان اور 
ما حکرنے پرقادد ہواوراگرمرد بوڑھاہوتو اس کےع مم نشجوت کا معیار ہہ ہےکخوائٹش کے وقت ال کےقلب می لم کت پیا 

و جائۓے اگ پل سے ترک تن تی او راگ رقلب میں پیل ہے مرک ت مو ج یق ا خ١‏ شی میں ذیادی ہو جا ادرگورت کے 















[فیوضات رضویه (ملٹغم) ط4 
لے اس ہرد کے لے جن س کا فصو لکنا ہواء ہو تکامعیار یر ےکریتقلب میں خوائش پیداہوادر ا تھلکانے وظیرہ تی 
لزتًاً ال ماگ رخائٹ ور پیل سے مج دش اوراگر یہ پل ےمج چو اس ہش ذیادق ہوجائے اودہ با تٹوطدے 
کربردڈودت شی ےکا ایک وت کا ہو حومت خابت ہو نے کے ل ےکا ہو 
تد گانے یا پوس پل ویر سے جوقرمت ثابت وتی ے اس ہی ریش رہ اور ردرئی ےکر اغزال نہ ہداگر ‏ اح لگانے یا 
میا رف د یٹ کے وق افزال ہوگیحرمت مسا رت فا تس گی کیوگہ اب اتزال ہونے سے ہے بات فاہت ہد 
جا ےگ کیو ناد یرہ جمار سک کا سب یل منا۔ اک کی مردنےہعور کی مقعدکی طرف د ھا ال سےقرمت ٹابرت یں ہوگی ٠‏ 
ار ںارک مردنےعورت کے پچ ےکی طرف بل کی عرمت ٹاہ یں ہوگی۔اہی ےہ اگرمردکےساتھ جا کےاقعال 
ےو مم ت ٹاہ ت کی ۷وی . اد 
۱ ا کی مردنے اپ وگ کے ساتھقرمت مصاہر تک تر ارکی اکا انتبارکیا ا ےگا اوران دفو ل شقن میاں دئی ک 
ددمیانئیحدلی ادگ جا ےکر اگرم دا تیٹل زادگ طر فرص تکافید تکرےبشنی دی ے ہیں کی 
نے ےئا ںکرنے سے پپییش ہا مال سے جتا نکی ھا تا کی بات کا بارکی ا یاودددنوں نیس جدائ کرای جاے 
گیائن ان عور تکاپدا ہر( جرثاغ کے دق ت٣ف؛ن‏ براق) واجب ہوگا عمق واج نیش ہوگا اوراس اقرار کے لے براوصتٴ 
شر یی تصرف ایک مرب اق رارکرلینا کاٹ ہے ہار اراقر اکر ضزوزیئیس ١ای‏ لئ اگرکوئی شف ان اقر ار سے رجر 
کر لے بین ایک مرج ا قرارکرنے کے بعد راکرد سے 3و ا نوا کو لئ کر ےکا ںآگراس نے وائعے مل اقرار 
کیاتھا تق عنداشددہگورت ا لک بیوئی ار ےک اگر چرامر انا ض گی جدا یکرادرےگا_ ۱ 
ا ینعی نے ایک ور ت کے بارے یلیر رضای ماں ے( مق اس کورت نے مج دددھ پلایاے) اور 
ار ہوک رص ہد جب ال کورت سے کا کناچا ہےاوری کر نے یف اھ کہ رف رئیا رضاگی مال تو ال صورت 
ساس کے لئ اس ثورت سے ہیا اکنا ا تنا جاتھووگاں ا ۱ سس 
یئ نےعورتکابو درب رکٹ ہیوت کے ماش ھاا ود کرچواد ا لک شرہگا رف ھا ۱ 
ا رکماکہ ریقوت کے س ایس تات پوس لی ےکی صورت می تو فو احرم تہ کاکم اکا دی جا گاج بک ککہ یہیشن ضہ ہو جا ۓکہ 
نے دق وت کے ات وی لھا وردوسرکی دوفو صودتقوں لمت امرف الگ دا گاب ہی لقن ہو جا ےک ے 
وت کے ماتحدمرزدہوئی ہاو عرم تک اعم لا پا ےگا اود پفرق ال وج سے خکہ اوس عامطود رشووت کے ساتھلیا یا 
ہاور پوس ذیادی شہوت پ ہو سے خلاف کیو نے اوزد دی ک ےک ہب دوفو لبڈ وت ےکی سرزدہوتے یگ رط 
ال صودت یں ہ کہ ج بکنٹرنکاء کے علاو وی او رض وک جوا ہواوراگ میٹ نے عور تک شرمگاوکچھواہواو پگ رکا کے 
شدت کے اتی ق سی صورت می ا کی باتک ا بای کیا جنگ ۔ کر یٹس نے عور کی این او رکا کہ : 


سے۔_۔۔_ __ _ _ےپع یر .۔ ے ‏ کے ہے 









[ فیوضات رضویه (ہلك) 
شودت کے سای ہی زا کی بات اتا ری کیا جا ےگاای طرعگورت کے ساتھ فدہ سواہا تا ای کی 
تم ہےےکہ ہا اکور تکی یقت رید ہوکر در اکوارکیااوکارلس و تشد تا ا کی بات ابا رکا جا ےگا۔ 
یٹ نے لوگوں کےسان اقرارکیا کیل نے فلاںعور تکرش وت کے سات ہوا یا لابو لا ے اون لوگوں 
نے ایس کے اس اقرا ارگ یگواہی دک زا سک یگواہی قو لک جائۓےگ ادرترمت مھا رت خابت ہو جا ےگ امیط راک روا یل 
ہلان نے خلاں کور تکشووت کےساتھ تیالو ۔کیاتھاقذا نک اگواحی ال جا ۓگ کیک شھوت ایک ایی چزے 
جوئی ایم معلوم ہوجانی ہے چنا خرن لوگوں کےحضو می مرکت ہولی ہے الکو دوک راو جن کیو میس کر ٹنیس ہہوئی ان کے 
باارے میں دوس رئیا علامتول سے ہت کامعلوم ہوم اکن ہتاہے۔ 
بے ہنی فی لکچونے ون ےکی حرمت مصاہرتکابیان : 
اض یی سحدی خر مات ہی ںک راگ رنش یی مدہیش کی نے ا نیل یکو کراب برن سے لپٹایااودال کا ہو لیا اد چھر 
جب اس سے جما کر نے کااراد کیا لڑکی ن ےکا اکیش تار لکی ہوںء ینکر لنٹ نےلیکوچوڑریا ا مور 
پیلک ماں یی نٹ کی بیو اس کے لے تر مو جا ےگیا۔ 
گیٹ سے پوپچھا گیا کرت نے اپ سا کے سادکیاکاہے؟ ای نے جواب می کہا کم نے جا عکیاے اذ ال 
صورت م بھی ترمت مصاہرت ثابت ہوا ےگ اگ چسوا لکرنے وانے نے رای می سوا کیا ہواودا پش ن بھی راہ 
.ذراقی ای جواب دا ورای کے بعد وٹ لاک کک می نے ہہیا تخل دی ا کا اقب از لکیاجایا۔ 
کیٹ نےکسی ای لونڈڑی کے پارے میں جوا کی یت ٹس بوىیکہاک یش نے ال لو کاے جم کیا ار وہ 
نیا کے کے لے لایس ہوگی اورگراس نی ایی وکیا کے پارے بیس جوا کی کی مشش ہے بی اورک 
ہے یکہاکی نے ال سے جا اق ال صورت یں اس کیل کے کے لئ میا ئزہوگاکراپے یا پک ال با ت کا اقبار 
کے ادا لوکیکواتیکلیت یس نےکر سے جا عحکر نے اوداک ریش کواپے با پکی میراٹ می کول لو یذ وہ 
کے جما مکرمکماہے جبک کک لقن کے ساتحد لوم نج جا کہ اپ نے ای لو کیاکے ات تما کیا ہے- 
اگ ری نے میاورت سےا شرط شا یک اک دہ اکر یلین شادی کے بعد شب ال سے جا کن ےکاارادہکیا 
معلوم ہوا روہ اکم ونس ہے پگ راس نےعورت سے پوسچھاکرتہاراردوپکار ہصرع زال ہوا ہے( مج یتھہاارے سرات سی 
ھردنے جا گیاے؟) عودستانے جواب د یہار باپ نے اس صورت یش آگر ٹس خاوقدای اک بات کااتتبارکر ےق 
ما شر ہو جائیگا ۔اورگورت م ری حایس ہوگی اور اگر دسا کی جات کااخقبا زرکرے اور یتم جھوٹ لی ہو اح 
ای۔٠‏ 
اک سی عورت نے اپے شوہ رک ےل کے کے پارے می کہاک را نے جیشہوت کے سا جوا ہب لہذ ایس اپ شوہ ری 











فیرضات رضویه (جلہم) ۔ 0 ] تشریحات عدايه 

یو نیس رت حور تکا ا بات یکا بارش لکیاجان ےگا بش ہ رکےلڑ کےکاقول مم رہوگ : 
ف رکشت ےرا کاراب نے پا ناک و کاو نب : 

ز پر تی پوسلیااورٹ پر ےکا کہ لگ ہووت کے اڈ اش ہرک باتکااقیارکیاجاےگادرمیاککا بد گار جک ان گر 

و ہرنے اس با تکچ۱لی مکرل کہ پوس لیا وت شہوت کی کے ساوت گردوٹوں میاں بیوئی> رجش جدائی ہو جا ۓگ ادیش ہر4 

مہرداجب ؟ہوگانگشو ہردوػأ جوا نے رش اذاکی ہا یئن سے صو لکرنےگا ج سک وج سے بیصورت حال پیداہوث نے 

کےا نے نیل نے کے لئ بتکم تکی ہواوراگر یترک فت ھی نے کے تقتصید ےی انی نو پک ری دصو لک رن ےکا 

نیس موا مسر ہر سر شس ا سا 

اس صورت یش پر ریش دی ہوکی نل سی طر بھی وصسو لی ںکرکتا کیو اح دانے ہعدداجپ ہوا دشایلے 

یی حد کے س اتکی مالی جرماندواج بجی ہوتا۔ 


ندکی ‏ ۓتحلققرمت مصاہر تکیفتی جز ات 

می ۶ 2 دو تر کی باندیی کے ساتح نا کیا ادد پچ راس کہا لک نماوند جا عکرتا با نکیا نے شوہ رکے 
لڑ ک ےکاشہوت کے ساتھ بوس دا اون نے دوک یک یاکمی رما نے میرےلڑ کےکا لوس شدیت کےساتھولیا ےگھر باندکی کے؟ ا 
ن ےکہاکہ یفلط ے؛ ا صدرت یما حع ضت ہوچائیگاکیونگیشہرنے اس جات کا اتارک لیا ےک ھی ری بیدکی نے شہوت کے اھ 

ہو لاکن شب ری پودامرداج ٹنیس ہدگا گی صفمبرداجب ہوگاکیونگراس باندکاکے مالک نے ا کا با وا یا ال 

پارے می لو یکاقولممتجری ہوگا ریس نےشہوت کے سا بو لالہ امی راو دامبردد- 


کسی عورت نےلڑائی ھکڑے میں اپ دادا کا عضأی لیو ہا ریش نےشہوت کے رای اھ تق کی 





با تکاافقمازکیاجایگا۔ 


سس ماس اھ ات ج سی وہررے جاغناعام 

۱ ہوجاجایاہذاش چا ےکیلاقی دیدےاکرزوفلوق ند ےراشا دفول کے درخیان جداقگرارے) چا لے 

پیل اگرشوہرنے جا عکرل ات اس پزعدواج نیل ہگ خواو ال نے جمام شی بلا ہوک رج یکیابو با شی رشب ک کیا ہد۔ اگ سی 

٠ھ‏ نے ایکعورت ‏ ےقرامکار کی ای کو یھی لکیا یٹس ےےقرمت مضاہرت ناہت ہ جال سے جی ےھدنا دخ رذ او در 

ق کل نٹ اس نمور تکیلڑکیکاعحغ یرہ ےگا من ےکر کیاکی سیا حکرنا اس کے یں بمیش کے لے ترام نے 

اود یبا با تک ول ےکگرمت:ڑنا سے خابت و چالی ہے ادراےے تی اننام چچزوں ےکی ثابت ہو چالیٰ جن سے 
حرمت مصاہرت خابت ہولی سے جی نے کون وفی رہ 

اگریخلا زیدنے خائد: سے نیا کیا اود زی کےلڑ کے نے ( جوخالد کے پیٹ یش ہے ) الد وکی بی سے چوغالدہ 









فیوضنات رضویة (لمم) تشریحات عدایهٴ 


کے پیلمشدبرسے ہے) نیا حکرلیایاخالدہی ماں ہے نیا حکرلیات ا کو م نل ے- 

کیٹ نےف پنوس لیر کرای یو کے جا کین دیکھا جا ےگاکردءکیٹابار یک تھاادرمردسےفَتصول 
کوترار سو ہونے ےیل روک تھا تد ہکورت ما کے بعد کش ہر کے لئ جس نے اس طلاقی مفلظہ دید یی ) 
علال ہو جاے گی اوراگ اتاج سکی وجر ےا کےکف صن سکوترار ہل ٹیس بوری ھی تددحوزت اپن ش ہے 
لے علالییس ہہوگی .(ا وی حا کیک ہکتاب النکائ ءبیردت ) 

مطلقہ بد کی عرت کے دورائن ا کی بن سے نیا ںکاگ 
(وَڈا صَلَق مرن طف بَابن از رَجيٌ لع بغز لہ ان تروَعِأَحِْمَ لی تَقَییْ 

عِتنك4 رَفَالَالشَفمِىٌ رج اللهِن انث الله عْ طلاقِ بای از اث يَجُوْزْ 

لان اع الیکا الد ِموی وڈ کو لھا تم الیم بِالحْرَةتَجبُ 
الد ۔ 7 

۱ رنآ نگاع اڈولی ام گا ٹس آشگایہ گاللَقةوَالْمْج وَلرَاشِ وا الْقَطع حر 
عَمَدُے وَلِھڈا بَقِیٗ الب ء وَالْعَدُ لا يَجبْ عَلی ِشَارَة کاب الطدن وَعَلٰی تَا : 
کِتَاب الُْدودِ يَجبُٔ ری ايك قة َال فی عق ايك فبتعقَق الڑک َ وَلَميَرَِمُ 
فی حَق مَا دُكرنا فيَصِيْرُجَايگا ۔ 

رم 
کے 0:۵ 
شماد کہ ےتا اکور تکی عزت شیگز رجاۓ 
امام شال ف مات ہیں :ا :اگ رحدرت طلاق با نکی وج ے ہو یا تن لاق ںک ید ے مایا اکرنا جات ہوگا ینک نیا کی 
طور تفع ہوکیاہے اورقائع (لژنی طلاق لد رآ 7 کی وج :1 اکر وھ مم ت کا لم رے کے باوجوداس (کیل) 
وی کےا ات شب تک لوا اس پرعدواجب ہوگی- 
ادگ یکل مہ ہے : پہلا ا ائی قائ شا گا متعف متسو کہہے پا نک نے 
ر وکنا ےپست (فرا ہ مکرا) ہے ہچ کرنے وی جن (ین طلاق )نے اس کےلیینی ٹا کے پا لکوستا خوکردیاہے۔بچا بجر 
ہ ےکم(اگرو عدتگزارنے والیعورت کےساتمصحب تک لیا ہے ) ق اس کے لے قدباقی ر گی( یی ےمم تہ م 

















فیرضات رضویه ممم) 
ہو این )۔ جا کک حداتمنی بے کراب لاق یش موجودعبارت ےقذ طابت ہوا ہے :یہ داجب کیل وگ الب 
”کراب النددڈ کا عبارت سے میفارت ہوتا ہے: رواب ہو جائےگی۔ائ کی وجہىہ ہے حلت کے اعقبار سیت زان ہھ 
گی ہے تاس صورت می (د یکرنے سے )زنا تق وکا او( نیا کا جم اس چ ےن می من نی ہو جس اہم نے کر 
کیا جو اس اخقتار سے دو مد( سم سرت ست 
شر 


حفضرف ام صی پر شوہ سرد شوو نب ول ارڈی٥لی‏ اش لی د1 لہ کیا1 پیٹ اشعلی دآد 


کم مرکم نکی جاخبر ہمان ارہ ہیں؟ ین یریب نک طر فکیا کپ می علیہ“ لہ ال مکی رتدے؟) تی 
> اشعلےدآلہٗ وم نے فر اق م کا یاککروں؟ انہوں نے عن لکیاکہان سے اح کرلیں۔ یٹ نک پیل اشعلی دہ لِ نے 
ارشافرا گیا را بات فرش سے زیو انہوں نے کرش کی اس ےکم اتآ پ لیا لی لہ نل مکی 
یش ەل چنا زرل خائل ہ ےکک در رے کے ہہجائے می ریی ہن میرےساتح ھا کی کےکام میں حصہ دا رین جائۓے۔ 


آ پملی ال علیہ 1ل یل نے ارشاوفرایادومیرے داسلعلال اود جائڑئیں ہے ۔انبوں نے ع رت کیایارسول انی اشعلی دلہ ‏ 
لم ہکا کی اطلا لی ےکآ پیم اشعلی دہ لہ عم دردوبنت اممسلکواںکارش جج والے یں۔آ آ پک اشعلیدآلہ 7 


ٍ ضر لاک شک کر نے رے یئ لاہ یرے دسنطا لئ یھر 
جس یہی سو جچسھ ا ۲ 

زنر ضائی: جا ددم حدیٹٹم 1900) 
ایک ؟ نکی عدزت مین ددسرکی بین سے ئا کیائماعت مل اما 

جلامرابن رای علیالرح کھت ہیں حخرت عبید بھی رہائڈدتھالی مکچ ہی ںکہ :محاببکرا مکا بھی ریس اس 
راونا یں جس طر ںکرنپر ےئل چا( رکعتوں ) وریہ نکی عدت من دوسری' دیشک جا مدان 
پایاجاا۔ں 

نی زوجیت کےنھوت می سج ۶۳ یی‌ٔ00۳م 
لنٹ و کا اذا سے شادئکرنے می وین( یبن رم ا قری(7/ 9 -8ح ) 

ق جب برفا ہت ہکا کرائھیک دو پک دک جآ پ کےم شی ہونا اہ ےک لا وکرا کا اس پراجھا ںہ ےک یھی 
ٹس کے لےے ی او کہ پارے زیہ تا زگ یئ ایک ہی وقت میں دوسب اس کے کا می ہوں ا کی 
وی مندج زی حد یٹ میں چھ یق ے۔ کر اٹ 

حقرت ناکم رر رت ے ےر ہے 














فیوضات رضویه (دمم) 


کاو ہایس ان ےہ ائویسلان ہی ریہ ٘لم سے اس ےگم دی اک ان و 
کرنے)۔ 
( زی یٹ( )٥198‏ 


ہمندرجہ پالاسلورسے ہوائع ہواکرمرد کے لیے یہ چائزی سکرو طلاق بیشن کی حالت مس پا نچ یا سے شماد کے ۱ال 
یکسا طر کی نے پان عودق کو کردیا۔ 

حا برگرام اورآ راع اورسمارے ال سفت علا کر مک وٹ اور ماع ےک ابی مرد کے لیے اپتے ناش 
ار ہیدیوں ےک بادورکھنا جا ئزیں بصرف نیک ری می اللرعلی یلم اس ہے تی ہیں دہ قر بد 04ء 


انی ریاظلام کےساتدنیا نکر ےکاعدن جواز 


هولايَسَرَوَغ الْمَوْلی آَتَة ولَالْمَراهُعَبْکَھَا .و الیْگاع مَا شرع لا مُعْمِرَاتَمَرَاتٍ. 





مُشَْرَكَنَيْنَ الْمَمَائِعیْنٍ ء وَالْمَْثُرْ يد فی المَالِكة فََمَیع وقُرْعٌ الکرَةَ لی 
انکر ۔ 
رم 





آ ا کنیٹ کے ساتحد یاعورت اپنے فلا کے سا تح شادی ئا سکر سے ۔ائ کی وجہ یہ ے کا کش رو ئا ۸ 802 یاے 
تاکم دہ ال تمرا تکوساٹے لاۓ جوڈکا حکرنے والوں کے درمیا شترک ہو تے ہیں او یم وک یت" نگ ہونے کےمناکی کے 
ا انار شر اک تک اد پش را تکاتصول لکن ہو چا ۓےگا۔ 

شمں‌ : 

حخرت رہ بن خابت سے روایت ہےکبرسول الڈپس٥لی‏ ال علی 1ل مم نے فربایا جس لاوق مت کے دن پرائمان ۱ 
رکتا ودواپنا پا دذسر ےک اولا وکونہ پل ۓ لی جوکور تک اورے ماملہہو(لونڈی) اورای ے ا ےن برا اس ےت 
نرکرے۔ بعد مشش ےاورگی منروں سے روخ بن خابت بی سےمنقول ہے ایل مکااسی پل ےدہفرماتے ہی ںک یکر 
شأف سی باند یکوحالہرہوتے ہد ےخریدرےذ پچ دا ہون تک اس سے جمارم ذکرنے ا باب میں اپودداء رپا بن 
اریہ ادرایسعیدرےگجھی ردایت ہے۔( جائع تر بری: جلدال: عدیٹ یمر 1135) 

آ زاؤگودقاں سے میا اودکنیٹروں ےج نشی دجام 

نلم مَسْمَطعنكُمْ وا لج الْمْحصَتِ الْمؤمنتِ ین گا تلگٹ اْعَاكُم مُنْ 

قََيُْمُ الْمُزّیتِ وَالله عنم باْمَأيکُمْ بَعَصْکُمْ مُنْ ن بَغْضِ فَالَكعُوْهُنَ با تِ آمْلهِنَ 


کٗچحٗحَُٗ‫ک_ِ‫ک_‪|‫|ھ](ٹ,؛|[(پ(_|‪وچپجک۱‪۔ےےے(۱۔ج(کککووپوریکی_پکجج--بجحیعووت:-ے لس ت 








[ فیں ضات رضویه (ِلڈ) 
اه اُمُوْرَهْیَبِالمَمْرُزْفِ عم 
وف اَمَو لٹ کاعلی امْصَتِیوَالفابِ ِِكَلِکن 

عَيٍٗ ال ينكُم وَآغ تَشيرا عَْزّلَكُمْ وَالل رر ,(انساء ٣۵‏ ' 
اورقم یر بے مقدودکی کے جا اشن کے ماج می آ زاوگو رج ایمان والیاں شہوں ت اکن سے نیا حکرے چچتہارے 
اتیک یں یمان دا یکن ری ول ہار ےایانکذب جانا یم ایک دوسرے سے نان سےا کر رگ 

کو ںکیباجازت سے اورتسب ضتورآن کے مپرآئس دوقیہی ش1 تں :رق لال اورنہیا نال ۔جب دہقیی 1آ جانمیں- 

اکا مگ یت انا پر اک خزاک یآ دشا ہے وأ زاگوقوں ہہ ہے۔ ىہ ال کے لئ تم سے نا کایشانفرنا 

تہارنے لئ ہت ہے۔ اورائنٹے دلاءہ ران ہے۔کنزالا یمان ) 

آززاؤڈودنز کی وسعمت نرک وا ل ےکا با یں سے اح کر 

حافوائ نکی رش کی ہیں ۔ارشمادہوتا ےکر ے1 زازسل ران گول اح اکر کی دخت وقدرت نہذ ربچ 








٠ مات ہیں طول سے مزا قد دخوائُل یی لونڈبی ہے ایا کی خوائنل‎ ٠ 


ان ج نے اق لکو واروکر کے پل راے خوددی توڑ دا ے؛ مطلب ہک راریے عالات یل مسلمانو کی لیت ٹیل جچھ 
لونڈیاں ہیں ان ے دہ ناب رش :تا کاو ںک یقت ای پان ے تم طک مرف اناد یکن ہوم سب 
آ زادادرففام رای رش یس ایک ہویلونکیکادلی ا کا داد ےا لک ا جات کے انی را کا شا نٹ ہوکتاءامی رح 
لا می اپن درگ ضا مگ حاصل کےافرا انا لیا نمی لکریکیل 

حدیٹ یل ہے جوفلاماخیراپےآ اکا جازت کے انا نکر نے وذ ہے ہل 7 کی ما کوک عورت جو 
ا لک اجازت سے اس لوٹ یکا لا دوکراۓے جوثور تکانیا کرک ے؛کینکرحد یٹ مس ےکور تگورتکا لیا شکراۓے 
کرت انا لگا عکرانۓے +دوگورقیں نا کا ہیں جواپنا ا ںآ پکرکی ہیں ۔ رف ایا گودقوں کے خوش دلی سے دے دیاکروگھڑا 
کرگمکر سنارف پہ اکرلوٹڈ یب ےکرک یک کے :درف راتا ےکر دا کرد گور بدکارقکی شرف ازخودرال ضہول :نہ 
ایی ہویں 1گکرکوئ ان کی رف انل ہوم ھک جا ای ہش دق علام یز اکا ہوں نیہ دگردار ول کہ او ھرادھآ رآ نایا ںکرل 
رکی اورپ چاپ دوس تآ خیاباتی چرس : جوالگی ہاور ہوں ان ےنا کر انی خر ۴ا 

ا نک دو یقرت ابی ے ایا ےکردوفو لکام تم ایک کی ہے یہاں احصان سے مراداسلام ہے یا یا دلی 
بد جانا ہےءابن ای حا ما ایک مرف حدیث میس ہ ےکا نکاا ان اسلام او رکفت این بعد یمحر ہے ال می معف 
ھی ہے اور ایک راو یکا نمس ای حدیٹ مجت کے لی وق دوسراقول شی احصاان سے مایا ہے رت ان 











فیو ضات رضویه ( كم) 
حا ساپک رہطا وس سعیدین جن قادہدخی رکا یی قول ے٠‏ 
انی کہ ہن ےگنن یمن 
امام لی رت ال علیہ ےکی اط رین ان کناب الیفائ می ماخ لکیا ہے ہٹیافرماتے ہی ںوی کانن گار 
ہج ےکد ہیآ اد کے کا می گی جائے +اسی رہ اما احصان یی ےکآ زاۂلمرے ما حر نے ؛ این عای سے 
بھی یمنتقول ےئُیی او بھی بی ککتے ہیں ہیی گکہانیا ےکران دوفوں ٹرآ قوں کے اققبار مع ھی بدل جات ہیں, 
نین سے مرا مکاح ہے اورانسن سے مراداسلام ہے 
امامان ج رمیا یکو پیندفرماتے ہیں ہشن اظاہرمراد یہاں فا کر دا لم ٤ہی‏ لے ہیا قآیا تک لات ائ پر 
ےےء اما نکا ذکرونقوں مل موجودہے بر دجصورت جمو کے رہب کے مطا ق1 یت کےسعنی می بھی اشکال باتی ہے اس لیے 
رھد اقول ےرلوڈیکزنا ایابھے پا یکیڑے ال جا یں مے نوا وو مہہ با کافرہہوشادی شدویاخیرشادیشدہ 
جو ہاو جود یکا یت کےٹشبد کا تقاضاہ ےکن حاون دی ضہہد ہیی ال کےلتاف جوابات د ےئ ہیں7 ہورکاتول 
ےک ینگ "جو ولاگیا "موم قد ےا لے ہے ان عامعاد ون یوعد بارےکامان یا یآ ت٠‏ 
کے لوم یرمق مکیاء 1 
ان یوں برحرقائ مکرنے مھ یپفبی اختاف واتتا ف استقد لا لکابیان 
: ً کرک رینم ہج ےپ لم روڈ دی تک وا دواد 
ہوں رسول اڈ زیسکی ال علیہ ھرنے جا بی نکی کے ابع مار ےگوف ایا چوک دہفقاس مرپھی اس لے جھے ڈر زا ہیں عد 
کےکیڑے کے سے بیمرضہجاۓ چنا نیرٹ نے اس وقت ا سے حد شہلگاکی او رض ور کی اش علیہ یمک خدنت داقیا نات 
آ پپانےف ایام نے اپچاکیاجب کک ولیک تھاک نہ ہو جائۓ عدشہمارناء 
مندادبش ہ ےکآ پ نے فرمایا جب بینقال سے ار ہو2 اس پا لکوڑے لگاا رت الو روف مات ہیں ٹل 
نے حضورسلی علیہ لم سے سنافرماتۓ تے جبتم میں ےکس یکیو کی زہکرےاورزنا اہ رہوجاے تو اسے دوعہمارےاوز 
ہا لا نہ کیج پا راگردو باروز کر ےت بھی عدلقا ے اورڈانٹ چک خکرے ئل راگ تس کی م رہز راودا ہر ہو اس ہی 
ڈالےاگر اک ری کککڑےکے بد نےعی ہو:ا و سکم می ہک جب ون با یل ای ےمرزد وی وف وش تکھ 
ڈانۓء 
بدا ین عیاش بن ابود ہی ٹم و فرباتے میں ہم چنرقرلی فو جوانو ںکوضرترفاردق شی ا تعلی نے ادارت 
گیالونڈیوں ےکن ایک بعد جار کر نےکوف بای ہم نے یں ذ ناک دش پچاس پچ ںکوڑےلگا ئے دوسراجواب ا نکاہے جو 















ا٦فدضات‏ ط : ۱ 
[ فیوضات رضویہ (جلٹم) بڑھاا تشریحات مدايه ( 


اس باتک طرف ےی کروی پراہضان یئ ویش وف ماتے فی کی مرا صرف اطوراد بھانے اور پاز نے کے ہے+ 
بن عباس ای طرف گے یں طا کس ستیدای وید داد ہرک یکا خر بکچھی بجی ہے ا نکی بئی داثل“ فبومآ یت ہے اوریشرڑے 
ممپوموں می سے ہے اوداکش کے نز ویک رین شتہ ہے اس لے ان کے ناد ک ای ککموم پرعقدم ہودنا ہے اودالو ہریرواورزیھ 
بن خالدکی حعد یٹ جس یل ہے ک1 تحضررت س٥‏ ال علیہ یلم سے پو پچ گی“ اک جب لوڈ کی زمکرےاورووحصن تہ ول ا لکا 
ا نہاواہوقکیاجائے ؟ آپ نے فر مایا اگوہ ہر ےت اے مزا پھرز 1 کر ےت پگ رکوڑ ےگا بے ڈالوگوایک ری کے 
گڑنهےبتہ قکیں دبچاپڑے ۱ 

راوگی حد بیث ائکن شاب فرماتے خی نکیل جات اترک مر کے بعد ہیف مایا شی مر کے بعد بی یں حدیٹ کے 


پت 


ماق دہ اب دسیت ہی ںکردیھ یبا نکی حدک مقدارادکیڈد ںک تداددا یش خر الج ےک کے بارے می ماف نر 


دیاہ او رج ےک رآن می مق رطوربرف ربا اگیاک ینا تک خبدت لصف عدان پہ ہے لی لآ یت دعدیٹ میں اس ط یق * 


درناداجب +واداڈ لم سای ےجا زیادوراحت لی دوردایت ہے جوسعید بی ضورنے بروایت ابع رپ لک نے 
صولانڈس نعل ڑل نے فا یلیڈ رشن ج بک ککہدداحصان دای ضہ ہو جائے نشی ج بتک اذا ہدج ے 


یں جب خاوندوالی مع جاے تذل پآ حعد ہے نت ال حد کے جوا ادا دالیوں پر ہے:رحد یٹ اب نی میں ھی 
۱ ہن دوفر مات ہیں اس مرفو کنا خطا ہے بی وقوف ہ لیت رت این ھپ ال٤وّلے؛‏ ۱ 


خیش بھی ردایت ہے اور پکا یگ بجی فیصل ہے اورسکیتے ای ںک رت کی اورفر تہ دای عدیشی ں ایک دا کا 
قل ین ؛ادرخخرت الد ہریر ودای حد یٹ ددسرے وا یکا پیل یں اورتحخرت ابو ہررودای خدبیث ک گج ی ان جوابات ہیں ایک 
سیک یکول ہے اس لوڈی پر جو شادی شدہہوال ران دوفوں اعادیث م۲ رہق اور اتی ہے دوسرے یکا عدیٹ 
لخط مکی رای یکادائ کیا واے اودرا کی دینل جوا بکافر ےہ : : 

تیسراجواب بی ہ ےکہ بعد یٹ دومجایو ںک بیےادرووحد شر ف ایک مھا کی ہے اورایک والی بر دودالی مقدم ے۔ اور 
تر یبعدیٹضای می بھی مروکی ہاو لی شرط پا لک سد ےک تخت عباد نیم ان سے جو بدری والی تھے 
ردای کرت ہی کہ رسول اڈ ی٥ی‏ الل علیہ یلم نے فربایا کہ جصی ۰ون زی کرےذ ا ےکوڑے اگ وجب ز کر ےت 
کوڑے مارد پھر جب ز اکر ےا کوڑ ےگ پر جب کر ےت دداگر ایک یڑ ےکے بد لے ہیا بنا پڑے۔چھا 
قواب بے دک ینا بھنڑں کسی راوگ نے جلرگاعدخا لکرلیا و پالقتا کا اطلا یگ یاہواور این جلدوعدخا لکریا×یٴ 
نظ جدکااطلاق تاد جب کےطورپیسزاد نے برکردیا ہوجی ےکرلفاعدکااطلاقی ال مزا بش کیگیاہے جو پیا رز یکیو رکا ایک خوش 
مب ایاجس میں ای مچوٹی وٹ نی ٹس اوج ےکرفط دا طلق ا شف پیش کیا سے ضا نے اب و یکول 
لونک کے اتزنکیاجی بیو نے اس کے لئے ا لکردیاتھا عالکراےسوکوڑو نات ےکور پصرف ایک زا ہے 









ا[ فی ضات رضویه (جلاٌّم) 
کداامامد ویر سا فکاخال ہے۔ع نشی صرف ہہ ےککوارےکوسویڑےاورشادی شد ہو ےکو جم ۔ 
این مایروخی رو یں حضرتاسعیدبئ تی کافرمان کروی نے ج بک کا نی کیا ات نیہ ماداضدجائے وا کی اسنار 
تی ےکن تی دوہو سن ہیں ایک ق ررکہپالٹ مارای تہ جاۓ شرحدتہادر بقل بالل خریب ےکن ہا یت کے 
الفاظ ہنظرکر سے یذ اد دی ہوادرعد یٹ ش کی ہو دوس رۓے“ یی ہیں کرعد کور پرنہ ماراجاۓے اکر یپوی مراد لے جائمیں 
قزاس کےخلا فی سک اورکوئ یم زاکی جاۓء 
پل ب یقاس حفرت ان عپاس دخیبرہ کےفے کے مطا اق ہوا ےگا۔ الد الم .را جواب بے ہ ےکآ مت می دلالت 
ےکیشحت لوک بر بذہعت؟ زادگورت کہ شی حد ہے منانحصتہہونے سے پی ےکتاب ونت کےموم مل ہیا شال ےکہ 
ا ےی سوکوڑے مارے جا میں بیس اتارک وقال یکافر ان ے(آییت الزانیده والزائی فاجلدوا کل واحد منھما 
سائصہ جلدق مز کارگورت زن کارم کو برای ککس سو کوڑے مارداویے محدیثٹ می ہچ تضویسلی ا علیہ یل فریاتے ہیں 
یر بات لےلومی ری با تمولوالل نے اع کے لئے راست کال لیا گر دوفوں جاخب خی رشمادی شدہ ہیں نو سوکوڑ ے اورایک سال 
: گی جلاؤلنی اوراگردونو ںطرفشادی شدہ ہیں سووڑ ےاورپچھروں سےد جم مکردینا۔ بعد 0 سکرشر یف کی ے۔ 
اورا یر عکی اور حر شی ںبھی نویں ؛حعضرت ادج نگ اہر یکا بیقول مان تخت شیف ہے ال لے کا شقلٰ 
نے محنہلون یو ںکو شتآ زادک دھھےکوڑے مار نےکاعذاب بیالن فر ایا" پا ںکوڑ ےت مرج بتک دہنحمتہ نہ ہول 
اس ےب زیادوم ای مزاداردہ کے ہوک خیں؟ عالائکہقاعدوش لوت ىہ ےکراحصان سے پک مزا ہے اوراحصہان کے حر 
زیادہزا ےرا کے ہن س کت ہکا ؟ ٰ 
خی رشمادی شدوبا دی یکی مزا لکوڑو لکامیان 
دشار علیالسلا م ے؟ پ کے مھار فی رشادئی شد ولو کی کے کی مزا ھت یں اود پ ایل جواب دنے ہی ںک 
اس ےکوڈڑے مارشکن پیل فرما ےکم ایک سوکوڑے لگا یل 1گ راس اعم دتی ہوتا جو دا دی ہی تو اسے بیا نکر ینا حضو رس 
علیہ ریلم پر واجب تھا ال ل کہا نکا سوا نے صرف ای وج ے تھا کرلون کی کے شادی شدہ ہو جانے کے بعدال ۓکوڑے 
مار کا بنا ورتہاس قی کے لگان ےک کیا ضرور تی یک ہسوالل می س کچھ دو ٹیر شمادکی شد و ےکیوکہپگ ر2 شادی شدواورٹیم 
شادکی شد و کوک فرقی می ضہر اکر یآ یت ای ہوئی ن ہوئی مجن چان دددں صددقرں مس سے ای کا لم انیس ہو چک تا 
اس لے دوس رک کی بات سوا لکیااو حضویسی علیہ نیلم ےآ پ پردرود پٹ کت لو چھا تپ نے اسے میا ٹایااور 
فرایا ملا ای رس ےج رات خودجاننے ہد:ادایک ردایت ہش ےک جب اشقا کا ران(آیت یا ایھا الذین 
اسنوا صدواعلیه وسلموا نسلییما) نازل بوااودسلوۃوسلامآ پ پر یکا ال تھاکی نگم د مال اٹ ےک اک لا کا 


یق اورانس کے الا وق میں معلوم ہیں صلو ک یکیفیت یا فراے- 7 












فیوضات رضویه (طلامث) 
ںٹھیک ابی ط رح بیسوالی ہےمفپو مآ یت کا تھا جواب ابوڈ رکا سے جوداؤدکے جواب سے زیادولدداے دوفرماتے میں 
جب لوت یاں شا دی شدہ ہو چا یتو ا نیز ا کادکیکی عدان پآ ڑھی ہے اس حدکی جوشادی شمد ہآ زادگودت کی ز تا کیاریکی عد 
اہر ہ ےک یآ اود کی عدائصودت مرجم ہےادر اگ ظا ہر ہ ریم1 اننس بسک تل یکواںصورت مل رج مکر: 
پڑےگاادرشادٹی سے پیل اے پا سکوڑےگییں گے کیولہاس حالت خ ل٣‏ توف یت کا 
مطل بکن مل ئل سے فطا ہوک اراس میں جمو کا یئاف ے_ “ 
ا ندم کی عدٹرنٹی اہب ارہ . 
امام شال رم تالل خی تذفرباتے ! ںکسی مسلرانکااس می اختلاف ہیی ںکیملول ہ ز۴ کی سزا رم ہے یئیس راس 
ےک بی تک ولا تک نل ہ ےکالن پ ینا تکاتصف عذاب سے او رحصنات کے لف یں جوالف لام ہےدہ گی دکا ہیدہ 
محسزامت ن کا ہا نآ یت کرد ے(آیست ان یضکح المحصدات) ملگز ر چگاےادر اضر فآ زاگورتّل 
ہیں اس دوقت یبا لآ زادشودا کا ایا کے مت کی ٹس بٹ ہہ ےک پگ رآ گ ےچ لکرارشادہوتا ہکان رڈ تا کا رکا 
سز رر گی زان لوط یں بر ےو معلوم ہو ایالم زا کاذکر ہے جآ بھی مکی ہواوروہکوڑے ہی ںکیسو ےر ھے 
پپای رہ جاتیں گے ربمق مگ ابی مزا خی کے یئ ہگ ۔ 
منداصرشںل ہے الیک واقعہ ہے جو ابوڈ رکے نمرج بک پچدگ دی دکرتا ہاش ہ ےک فی لو یانے ایک فام ے 
زنا ار کی انراسی ز نا سے پچ ہوا جم اگوی زاین ےکی مقد منرت عثان کے پاش پہچاآ پ نے رت یکاہ کا تصفیہ 
سوا ضر ۰ی یچ ال عنہنے فر مایا یس دی فیص اکر و ںگا جوررسول ایل ال خلیہ یل مک ہے پا کا مچھا ہا ےگا جم سکی 
پیرلونڈئی ہے اودزا یکو پچھرارے چا امیس گے پچوران دوفو ںکو پا پا سںکوڑے لا ریگ اکہاگیا ےکمرایفوم ‏ ےکحیہز 
ہےاعلی کے ساتحد ادا رش جج بک دہ شا دک شر ہوں تو ان پر ہد تآ زادگودتقوں کے؟ گیا حد ہے یل ان پر دم مفصرے سے 
کسی صورت میں ہے انی نل از فیا نہ بحد ئا +ددفول عالتول نٹ صر فکوڑے :جن سکی دی حد یٹ ے:صاحب 
مصبائ بجی فر مات ہیں اورضرت !ما شا فی بھی ا یکوذک کر تے میں ٠‏ 
ایام لی اپ کاب لن دآ ار ھی اسے لا ۓ ہی ںان بقل لفظ ا یت سے بہت دور ہے ال رح کی سگادٹل 
صرفآیت ہے اس کے سوا چس ٹیس اس کے علادہ یآ داہو ا ع رح کچھ جا ۓگا؟ اور بی کہاگ یا ےک مطلب پیر ہے 
کیشادی شدہہون ےکی حالت می صرف امام تی حا مک رسک ےا کون یکا ا لک اس عال ماس پرعد جار یی لکرکتا۔ 
۷ ا رم الل علیہ کے رہب می ل ایک ول میا ہے ہاں شادکی سے چپ اس کے مان ککوحد ار یکر نے کااخقیار ہے بللہ 
م۴ یلین ددنوں صورقوں می حدآ گی دیاآ ڑگ رہ ےکی اود یی دودکی بات ہے ا ل ےکآ یت بی ا کی دلال یئل : 
اکراکر یت : ہون ق2 ہی جان سے تےکیلونڈ یوں کے بارے ںآ می حد ہے اور صورت می ای بھی موم می دال 









[ فیوضات رضویه (5ج) __ ("4 

کرک ےکوی عرش سوکوڈے اوران یی جار گکرواجب +دھانای ےکرعام راقو سے ثات ےہ 

نت بی شی اتکی عنہرے مردی سےکراوگواپے آجتوں بر خدمی ار کردشادی شدہ ہوں یا ٹی راد شواورر: . 
عیام حدیشیں جھ گی ہیں جن مس خاوروں وا اور اوندوں کے لیکو تی ل یں حفرت ابو پر ہکا ردایت وا 
حدیٹ ڈس ےس پورنے ول ) کلڑی ہے پر ےک جب ریش ےکوی ذ کرےاو برا لازنا ا جرہدجائے و اے 
جا ےکسا پڑعد جار کر ےاورڈائٹ ڈیٹ کرے( ھصس) 

فرش لوط یکیز کا لک حدی کن قول ہیں ات2 یک جب تک ا ایا بوااے پچ ںکوڑے مادے جائیی 
گے اورفیائ ہوجانے کے بعدیھی بی عدر ہ ےکی اوراسے جلاؤ نپ کیا چا؟ ےگا انیں؟ اس ین قوگی ہیں ایک رےکجلا نی 
ہوگی دوسرے کہ نمو تیسرے ےک جلا فی یس1 دسا لٹ فا رکھا جا گنی چرم ےکا دیس کل دا جا ےگا پرےہال 
کائیں ءپپراسالآ زاشودبں کے لے ےہ ییتنوں قول اما انی کے نہب مس ہیں٠‏ ۱ 

ام ینہ کےنز دک علاڈن ینز کے ود یر دہ دش سی امک راے یم مقوف ے اکر جا جلا اد بانہ 
دے دوورتہب اکا جم میں وافل ہیں۔ 

ام الک ےب می ہےک ولا صرفمردوں کے لے ود پچ اس لکل پش مرف ا سک اضاقت 

: ے لے ہے اوراگ گور تکوجلای نکاگیا و فاشٹ جس ےگل جا ےگ اومردوں پا عوقو کے ارے بش دی ٹکال ےکی 

دی صرف جخرت عبادداوزجفرت الو یرہ سے بی مردئی بک ضز صلی ال علہ یلم نے ا زانی کے بارے می جھ کی 
شرادکینیں ہولی عدمارنے اورک سائل دنس ناد ہے اف با یھ( فارگ ) ۱ ۱ 

ال سےمعی مرادمجی ےکا کی تفا تر ہے ادرگورتکوزگن سےا لے انے میس یفالت پالکل یئن ہکی دانڈر 
لم دوسا قول یہ ےکیلویکوائ نکا زا از پرشادکی کے بعد چپ لکوڑے مارے جایں کے اؤ راد بدکھا نے کےطور پہ 
اس پحمار ہیی جانےگائکن ا کک مقر ریس بیلےگز رکا ےک مدکی سے اسے ماراشہائ ےگا یےجرت سعید 
ب سج بکاقول پل ناگراس سے یراد جا ۓےکرمرے سے مھ مرن شہچا ہت ین تاویگی ہی ہوگی در قول ٹالی ئل 
اے دا ل کیا کا شی ےلٹادزے پل سوکوڑےاورشمادیی کے بعد پچا اس جیے کے دا ۶اقل ےاریتام ال دے ٰ 
داقول ہاور کشا سے پل پا کوڑےادرشادی کے بعد ربج کسیڈ کقول یلکن مق لچگاپوداہے۔ دنہ 
قاںمرعرب۔۔ ت ےت 

چرذربان ےک ویو سے یا عکر ان شر کی موجودگی نم ج بیان ہوٗیں ان کے لے نہیں نا یش وا ہو نے کا 
خطرہ ہواو تر داس پر ببت شاقگز رپا ہواورا لکی وجر ےضت لیف یش ہوق یلگ اسے پاک دا ندال سے لیا ںکرلیتا 
انز ہےگواس عالت می بھی انل سکورو کے یھنا اوران ےنتا شکرنا بہت پناس لے کال سے جواولاد گی ودال 















ہہ می نے 7 : 
فیوضات رضویه (طرتم) 4٦(‏ 


نہوگی ‏ رارق مب کرد تھارے لئے ال ہےاورا ڈو روریم ہے۔ 

نکی سے کا یش جمبورعلماء کے اتا یکابیان ۱ 
جمبودقلاءنے ا لآ یت سے استدلا کیا ےکاویڈی ے ا بائز یلین ىیاس وقت ج بآ زادگورفاں ے فا 
کرنے کی طاقت نہ وادر شی ر کے ےک طاقت بی از ناوات ہڑجان کا خوف ہو ۔کیونکہاس میں ایک خرال اق ہےکراولاد 
خلا شی جال ہے ددسرےایگک ط رح ہ ےکآ زاوقور تک ینوک رلونڈ یو ںکی طرف متوجہونا۔ ہاں بج ہور کےتخالف !یم ابوفیقہ 
اوران کےسائھی کے ہیں بردوفدں جات ش میس بلگل نس کے میا می سکوئ ی1 زاذکدرت نہ ہوا سے لونڈ کی سے کا از ہے دہ 
لویی خواو موم ہوخواداہ لکتاب نٹ سے ہو۔ چاہےاےآ زازثورت سے ا حر ےکی طافقتجگی ہو دا سے برک کیک توف 
۱ بھی نہہوءا لک بڑی :یل ری یت والمحصنات من الذین اوتوا الکتاب من قبلکم أ1 زاؤگورٹس ان ٹل ےھت 
سے چپ کاب الد گئے یو دہ مک میں یآ یت عام ےجس مآ زاواوری رآ ادس دی شال ہی اویصنات سے مرا 
ادا پا مت کو رت ہیں این لکنا ہرکی داللت بھی ای ملہ پہ ہے جدجسورکا رب ہے۔(تفیرای نکش رضا:۵٥)‏ 

بل کاب گورت کے سا تنا حر کامالنا ۱ 

ٰ ر رَجوز تَزریخ الکكبِيَتِ ) لِقَزلہ تعالی روَالمحْصَتات من اليْنَ رتو الكَتَاتَ 

۱ پان الْمَف انث ء زا رق یئ الکن ار ات عالی ما لت نفد ِن مَاء الله 


ےئ 





تید 
...ول کاب وتوں کے اتوشاد کر ا ہے کی دیل اتا کا یمان ہی .اوران مش سے پاکدانا ور 
نی سکاب دی ہے '۔(یہاں الس محصنات ہے مراد الد الک عگور٘ں ہیں ای کورت مش1 اداورکنی کے درمیا نل 
فر ٹیس ہوگا'جیاکیننقز یب اہ ا بارے یں یا نکی گے- 
مو عو ری ںکافی نمو 7 
وو تنفرفج من جرم لطر ای یکتاب :جا ابیا ں لعج لآیيالترآ نل المحصنةکتحریفب/رتے ؛دۓے کے 
یںد 
تحصن ء حصانةء اور حاصن من النساء 


ج کو ی عو رت عحذت ذلحصمت ایارک ے کیا جانا حصىتء 
۱ مدکی خفاق تکرنے وائی اور بے حیای سے 


رز می ےیور تعاس کہا یا اے ...سادا ترل بیگاسے :شرگا 


کے اک کےلوڈییاظلام وگ ہا گر انف ریب ووق ا کی ریا ولا دا کک تا کیکککیت امام شافی حول ق کے مطابق 








ا[ فیو ضات رضویه (مخ) 
نے دا یوک کہا جات ہے لی اکرانٹ تھا یکا ران‌ے ( ومریم ابنت عمران العی احصنت فرجھا ) اور رگید 
ران جشکی نے اتی نا مو کی تفاظ تکی۔ 

ای نے شک وش سے ابی طاق تک اور رو ہے حیائی سے اتپ ےآ پکود وکا ء چرس کے بعد صا تال نے منررج 
یگ فر مان باری تا کی کے ہار دش خقلف اقوالائ سی ہیں : 

( والمحصنات من المؤمنات والمحصنات من الذین أوتوا الکتاب من قبلکم ) اوروخول ٹل دے 
پاکاگو رت انیم یک لکتاب د یکن ےا نک پاکازنورش۔ 

ابن ہج یریک اکنا س ےکددوسرو ںکاکہنا ہ ےک راد تھای نے اپے ال فر مان سے میرم رادلیاے :( رمویوں میں ے 
اابازگور اورتیںق حث لکتاب :لگن ا نک ہاگ رش ) ٠‏ 

یی دوٹوں فرقوں سے اکا چاہے دہ تایآ زادورنش ہوں بالونڈیاں او تعالی نے اس قول یش سے ال لکتاب 
لوییاں جودیپن والی ہوں ان سے کا ںکرنا چان ہے اورسومنوں اورائ کاب یس سےےتراممىکار یکر نے دای موتں ترا مکی 
ہیں۔ 

راس کے بعدرص او تھالی نے ا قول پ ربکا یآ ئ لکرنے کے بعد یا یکا کہ :ا لتق رکامنددت ذیل فرمان کے 
عم می اخلاف ہے :( ونیم کک تاب د کک ےا نکی پاکیازگورتس پ کیا اعم عام ہے اکا ؟ 

ینس ری ن کاکہنا ہے :پان ٹس سے عفائکف کے بار وٹ عم ہے ؛کیونیحنات جی عخاکف ہیں اوران کے لیے پر 
ای لکنا بکی 1 زاداورلون کیا سے کا حکرنا از ہے چا ہے دوذمیہ ہو با گر ہے- 

اوداس می نہوں نے مندرجرڈی ‏ فر مان ای تھالی کےا ہرس دلی لک ہے :( او نیم یئ کاب دی ان 
کیا پک بازگورٹش ) یہاں برمھ عفاکف سے ڑم دوکوئ بھی ہہ دہ رق لمحصنات سے مفائکف مراد لیے والو کا ہے ۔ او بج 
دوس رےمفسم ری نک اکنا ہ کہ یہاں ے ا کا بکی دوئورقیں راو ہیں جومسلمانوں کے ذمہاورمعاصد و یٹ ہول لین جال 
حر بکتال یکی مو رٹ مسلمان پبترام ہیں۔ 

ان جر می رص ال تھا لیا ےکنا یگورت سے ڈیا می ایگ بہت بی امش رط ذکرکی ےجس پر ہ ملا نکوفور لک کر ضروری 
ہے جو فا کےلما تک مل ربتا ہواان ےشاد/ن چاہتا ہے دہ ال پرفو کر ےکہ :فا حکھرنے ولا ایی مک ہو چہاں پ 
اسےاپکی اولادکے بارروش لکف ری بجبور سے چان کا خدشہہہو۔(جائع البیا گن تادی لآیاتالقرآن( 8 / 165) 
یں سے بکا مک شی راہ بکامیان 

حافظای نیکی رڈشت ی کھت ہیں ا نکی ورقوں سے نا حکرنا اوران کے زع سے ہوتے جافو رکاکھانامنورح ہے۔ پال الوڈڈر 
ابراڈی ین خالگی جوشافی اورا کے ساقھیوں میس سے تھے+ اس کے خلاف ہیں ء جب انہوں نے اسے چائکبااودلوکوں شس 


ب.......--۔-۔.۔۔ےوےےےے۔ و وجوججو_۔ےجژج٦جکچپ]۰:]:-<‏ تحت رت 










فیوضات رضویه (جلٹم) ڑ۳ 
ا کی شہرت ہدک یت فا نے اس قو لک زبروستت دید ے- 
ہا کک یرت امام اھب نال نے قوف اک اڈ راس منلہ اہتنا مکیطر ہی ہش لکا با بنکن اہو 
ٹڈرنے ایک حد یٹ کےگم وکسا نے روک یق کی دیاہوٹس می ش عم ہک ہچوسیوں کے ساتھاب لکنا بکا ساط یقہ بت شین اوت 
بردایت الن الفاظ سے خابت یئل دوسرے بی ردایتہرگل ے+ 
الہ ہف شریف می رف انتا ےکج رک جوسیوں سے رسول ایی العلی لم نے جز یا علاہ ہن سب 
کے ہم کیچ ای کاڈ دکی شی لکردہ دی ٹکواگ رہم مان لیس بھی ہ مکہہ کت ہی ںکراس کےموم ےبھی ا سک بیت می کلم 
اتائیکورمل ناکرا کاب کےسوااورد بن والو ںکاذ یھی جوارے لے قرام مابت ہوا ہے ؛ بجر رماتا ےک یہاراذ یھی 
ہیارے لے عام ایت ہکا ہے پھر فربا تا ےکرتہاراذ چیا نکیل علالی ہے لت تر یں اپناذ یرکطا سے ہو۔ ہیا ارک خر ٠<‏ 
شی کان کے دن می ا نکیل تہاراذ ہچ رعلال ہے ال زبادو سے زیادو اتا اسکما ےکہیہائل با کی وکا چھی ان 
ک کاب شس میگ دیاگیا ےکر جالو رکا ہلل کے ا ہوا ہوا دوکھاسکن ‏ با ظا رس ےک رذ کرنے والا یں میں * 
سے بد یاان کے اگوی اور ہشن زیاددباوزن بات کی ی٤‏ ے_ ٠‏ ۱ 
فا کی اجازت ہ ےک ایل انا ہیلا وج کان کے ذ نے ہدے جائرت مکھا لت ہو۔ یکو یااول بی سطور “ 
پہ ہے :جس طرح حضوسلی ال لیب یلم نے عیدال ین الی بن لول ماف نکواپے خائ کرتے ہی ںکفن دیج سکی وہ سےکنخل 
جعفراتانے یمیا نکیا جک راکیان ےآ پٹ کے پچاہحفی تع اہ کو اکتادیاتھاججب دومد یٹ ل٢‏ ۓ ھپ نے ا لکا 
لہ چکادیا۔ ہا ایک حدیث یس ہ ےکن کے سوای اورک بھ فی شکراوراتاکھانا ہز رہ زگاروں کے او رلفیکو رکا ا ے 
ال بد لے کےخلاف نہچھنا ای ؛ تاس ےکحد بی ٹکایگمپیطورپیندیدگی اوراضلیت کے ہوہواڈئلم - 
رارزشاد ہوا کہ پک دایکنا من ع۔گوروں سے نیا حکرناتارے لئ عطا لکردیاگیا ہے بیبطورہیر کے ایا ے 
ایس کے بعدمی فا یق سے پ پیٹ نی ںکناب د گے ا نکی عفغنودقول ےی ا تی علال ہے رتو لچھ ہےکرٹرار 
محصنات ےآ زارگورتل ہںش'قلونڑیاں شہوں- 
ہت ریقل حفرت چا رک رف موب ہاو رمحضرت میا رکے الفاطنیہ ہی ںکیحصناتٰ ےآ رادعراد ہیں اورجب بی ےل ہہال 
اس تو ل کا وو مطلب لیا جاسکتا ےکلونڈیاں اس سے ماد یں دہال یعف یھی لے جاسکتے ہی کہ پاک دامن خذت شعار :کہ 
اٹہی سے دوسریی روایت ان دیلشوں میس موجود ہے :جم ہیی کچ ہیں اود ہیزیادلھی کی ہے .تاذ می ہونے کے اتی 
خی رغیفہ ہونا شائل ہوکر الیگ چی باعحٹ ضمادنربن جا اودا کا خاو ظصرف نمو ل ری ٤ور‏ پر برکیارائے پر پل پڑ ےیل 
با ہ ربچ ٹیک معلوم ہوتا ےک یحصنات سے مرا دعفت مآ ب اود برکارگی سے بپچا ول یاں جلپا ایل سے دوس رک یآ یت مس _ 
بحصنات کے سا تھی یت ر(غیر مسافحات ولا متخذی اخدان) آٍے۔ ء 

















فیوضات رضویه (جلیّم) 

علا اوس ری نکاس می بھی انتلاف ہ ےک کیا1 یت برا یع زفورت پش ے؟ خواود ہآ زارمینالینى ہر؟این 
ج یشیش مل فک ایک اعت سے ا ےق لکیاے ج کے ہی ںکیحصنات سے مرد اک داصنح ہے ؛ ایک قول بٹگ کہاگیا ےک 
ہاں مرادائ کاب سے اس راکورس ؟ ہیں ءامام شا یکامجی غروب ہےادد یگ کہاگیا ہےک رای سے مرادذہ یٹور میں 
مواۓآ آ زاوورتں کےاور دحل یآ یت ےح(قاتلوا الذین لا یومنون بالله ولا بالیوم الاخر) 2 ہلان لو جواٹر 
پراودقاصت کے دن پر اما نل لا تے ؛ چنا ینف تکبدانف کن رھ رام گول ے نیا حکرنا جاونئی جاتنے تھے اورفرباتے 
تھےال سے پڑاشر ککیاہوگا کرد تی ہوک را ںکار بجی نے اود جب رہش رکھب ری قوف تق رآ موجو دہ ےکآ یت( ولا 
تنکحوا المض رکات حتی یومن) ار ]نیش رکگورتقوں ےکا :کروج بک ککمددایمان ن لأل٠‏ : 

این الی عاتم مس ححضرت ابن عبال سے مردگی ہ ےک جب سش رکیگودرتوں سے ٹیا نرک ن ےکاعم انل ہوا صھا ہن سے 
رک یئ یہا لیت ک کہا کے بحدکیہ یت ا لکنا بک پادالننگورقوں ے کا رن ےکی رخسمت پازل ہوک صھاہرنے ال 
کتابپگورقوں سے یا کن او ھا ہک ایک جماعت سے ایلیا ئا ی؟ یتکودینل بتاک رکم نے خابت ہیں گویا یسور یقر 
1. بی تک مات میس برداخ لپھی لیکن دوسر ی1 یت نے ای ٹف کر دیا۔ یراس وفت جب ہہ مان لیا جات ۓےککماشت دا 
1 7 یت عم میس بیکی دا ل ٹیہ در قرائن دوفو لآ یتوں می سکوئی معا رش یی ؛ اس لن ۓےکادرٹی بہ تی1 توں یس عا عمش کین 
سے نیس الگ میا نکیا یا ہے7 مت لم یکن الذین کفروا ۔قل اللذین اونوا الکتاب والامین۔ بن رر ےجب 
) و ان کے مقردہہہردے دوووا پٹ کیپانے والیا اہول اوران ےرا اداکمر نے وانے ہوء 

ححقرتٰ جابر بن عبدایہ عا شی ابرا ہیی سن بضری کا فی ےج ب کیل نے سیائورت سے یا کیا اور رغول 
سے پپہ ال نے بکار یکذ میاں بیو تغل نکرادی جا گی ادرجومبرخاوند نے عور تکود ہا ہے اسے وا دای جات ےگا 
(ایع جریی) رف رما تا ہم بھی اک دان عفت مآ ب ہواورعطامی یا شید ہب رکا رنہ ہوڈ۔ بی ودتقں یج ظ رع پک داصن 
اودنیغہو ن ےکی ش رذگ یھی مردوں مم بھی بجی ش رط ذگائی اورساج بی ف با کرد ہ کھلہبدکا دنہ ہو ںک اوھ ادھرمنہمار تے کچھ رتے 
ہوں اورضہاییے ہو سک نا ٥لت‏ سے تر 1 کر یکرت ہوں. سور وا یٹ لپھی اس ک ےتا لھگ رچکاے۔ 

ححفرتامام اترام ی طرف جے ہی ںکہذامیگورتں ےوہ سے پیل ہرسی بھلآ دی یکونکا حکرن چان یں ماور ‏ مج یمان 
کے نز د یک مردو ںکابی ےک بدکارمردوںکا یا کی ککارفت شع رورقوں بھی تا چا ہے جب تکدہ پیا ضکگر بی اور 
اللمزبلکخل ے ازتاآ جایں ۔ا نکی دی ایک حد بی ٹچھی ےجس یس سےکوڑے گا یا ہواائٰ انی سے می نیا ںکرسکتا 
ہے فلیفیدال وشن ححضر تک رفاروقی نے ا اک مرجفرا کم اراد کر اہو ںک یلاک نکد کر ےمم اے وگڑکی 
مسلمان پاک دالنگورت سے نکاع شکر نے دوں اس پرحضریت الی ب نکعب نے عو کیک اے اع رال ون شرک اس سے 
بہت بڈاہ ال کے او جودجی ا کی رقول ہے۔اس رمآ یت زالزانی لا بنکح الا زائیتہ او م رکعہ ) ان ,کی 





. ی۔۔ں۔ں۔_ 








فیوضات رضویه (جلڈم 


) ج۵ تشریحات ھدايه ۱ 


رم دی ا دک ری مکالت وا کے ناض ارات تار ا ال ارت اود ووآخرت 
نصانیافنیںں ٠‏ 


. ہگ مب ا تنا با ئن سےعدمنا ںکایان 


عمبداملک بن مردان نے اپنے دوس تکوا ایک کوک ہرک پچلراسی سےا لوڈ یکا عال پا مھا ال نٹ ےکہامیراارادد ےکہ 
میں1 لو کیک ہکردو اپ مین رووا سے جا ]کر ےمیدالک ن ےکیاکہمردان تھ سے ذیاد بر ہی زگا تھا ئل نے 
اپن برا اہک ا کردا کے شی انکر نے ا سکیا پنڑ فیا ںگحی ہوئی گی 

کہا الک نے یرود لوٹ کی اوھ رای لونڈڑی سے یا ں کر درس تی اوراڈونل جلال نا تاب می جوائ لکنا کی 
شودٹں ےا درس گیا یاہے ال ےآ زاوگورس مراد ہیں اوران بل جلالہ نے فر مایا ج وش تم جس سے ما نآ زاوگورتں 
سے گا نکر ن ےکا طات نر تو دہمسلماانلونڈیوں سے نیا ںحکرے الد نے مان لوٹ یں ے نیا ح کر ناعلا لکیاے نک 
ا کا بک لوڈڑنوں ےالبد تہ یبودگی اھ رای لونڑیی ےار کے مال کک جما کر درست سیگرمش رکراونڈیے درس تل 
۔( موطا ام مالک : جلداول:حد یٹم 1019) 
ا اتا بگودقال سے کا کی اباجت کے اسباب 

اب نیم کے ہیں زف تن یکی تا ارت سے ا حکرن چان ہے ا بھانددقا یکاف ران ے: اود اکا نون 
رش :اوران لوو کی انکور جنہیںق ےن کاب دگیگنی ہے ) ہا ںحسنات سے مراد ادا ن کو رب ریس میں ہاور 
محصنات ائر مات شنل یکا ذک زور7 النماو یش ہوا ان سے مرادشھادکی شدوئورٹس ہیں + اور ایک قول ہیی ےکہ :نات 
مبائح ہیں دہ ذاوگو ٹیس ہیں1 تی لیے تا بکاڈی طلل ہس کن پہلا ایک دج ا تک ماب یباقو لگ ے پچ رای 
کے بدا تم نے ان دجو با تلاگی ذکرکیاے. 

تید کہا فان وتھالی نے جار ے لے ای کنا بکی کان او ارحفت دکصمر تن کی ماف ک مورک سیا کی ہیں ہاور 


ہارے نیس ایڈیم کےا ورام نے ای پگ لپ کیا نا شا نی اتال عد نے خر غورت ے ٹا دک کی ءاور 


رین خ ہیدان شی اتی عنرنےگھی ایک میسائیٰگورت سے شاد کی ادرھذ ینہ شی تھی عنرنے ایک ید کوٹ سے 
اد کی 
عبدا رین ات کت میں مائے اپاپ ےعافتیا امہ :الاڈ یائیسائی ای ودک کورت ےشادل 
مکنا ہے ؟انہوں نے جواب دیا: اپ رتا وگ درا یل سا کرام نےبھی ال پش لکیا 
ہے۔(ا ہام ال الزیۃ(2 /۔( 795 - 794) 












._ٌ-_-.ی..حوسےتپچپے._مےفبنب-ے-حح۔.::-ٔ:-ٔ ے<- 






[ فیرضات رضویه (ب) ٤ 4۳٣‏ 
رہم اس کے جوا ہیں کک دش د اتل اتا کن جماریاداۓ سے ہ کیا ایک امو دک تاپ 
مصلما نپ سکواس وقت اب لکنا بک عورت سے شا دن کرک جا : 
ا ینتا بک کورت سے شاو قکرن ےکی شرط ہےکردورتدخقت وص تک اکراود پا الکن وشن اس وقت ال 
ماشرنے اب لکنا بکیکو رت عفت دنعص تک ما لہ بن یم ہوگا 
اٹ کا بکیگورت ےشار ی کی شش شال ہےکرولایت وت لاٹ کوعاصلل ہن اس دوش جوعال 
ےرہ میک چٹ کا رد الک یں اکر اب کا بکائورت سے شاد تا ہنذدواے ا ںگورت سے اپ تو1 نین کے مطالق 
شادی کر نے کا اد درد مایا لہ کر تپ ےخلا ک جراج اوت 
ایاجاتاع۔. 
اور × دی ولا 2 بھی اعتراف نی سکر ےکہدہ ای بیوئی اود ہو لکاذمہ داراوران بر حاگ) ہوگاء یے سی 
عورت ناراش ہوئی تدگھرانہجاہ ہوجاتا ہے اوردوکورت اج تک کے قافو نکی طاقتت سے بچوںکو نےکر بی اتی ہےءاوراگر 
کفری لک می :بھی راتقی ہو پگ لان ملک می مل ہونۓ کے بعدیھی خزاوند ے نارپگی ہون ےکی صورت میں وہ اپ 
سفارت ان ےک حددے بیو ںکوہھین لی ہے+سلنان مات ککا ا نکفریییھا یک کے سان ےکور ہونا اورسغارت مائے کے 
سا نے نہک رسک ناکسی پرچھینفیکئیس ہے؛انالڈرواءالیداجعوان 
ن یکر ہسلی ال علیہ یلم نے ںی مسلمانگورقوں مس بھی دی نکا لت مکرنے والیعورت سے شاد یکر ن ےک ترغیب 
دلائی یکن الما قورت اللہک ت ح یک اٹ کے باوجوددین اورا خلا قکی اکلہ توق رسو لکرمیمسلی علیہ ریلم نے ایی 
عورت تاد کی تی فیس دا گی . کیونگیشا دی صرف مباشرت دجما واستقحاغکانام نیس ہے ؛ بلک شا دن ارڈ رجا وتعا 
اورماوند ےت کی دک بھا کا نام ہےءاورامیطرم خاوند ےگ راودا کی عمزت و ما لک فاظت اور کت بی تکوشاد 
کھاجا ا ہے :ا رای ککایگورت چو کی تز بی تم یر کرت ےک دو ارک اھطا عم تر یں چک دوخو دا کی اطاعج تال 
کرک اور شس د ینکر دوخ ڈییں مان ئن دن پاپ چو کت بی تکی ےک رجگ 
اور ناونداپے چو ںکوا می اں کےسا نے پچوڈد گا جوا کے ناتیشر ککر اود تال کے انرک پرے؟ 
الیے رہم شاری کے جواز کت بھی ینہ ا سکی میتی کرت ماود نی ال٠‏ یا خیب دلاتے ہیں٠‏ 
۱ کین ا سکااضجام اچھا یں بلہد انل وولش رک وانےسلرا خی کو اپ ےکد ودرک ےکہاپناخطف ہکا رکور اہ ےە اوران 
یپچوں کے رین اوران کے تق لکو نظ رھ سے سک یشہوت اوردنیا کی کا چوندر شی اندھا نکر دے ہرد ای صلحجت کَ 
خاطلر با ھا ہرک مال دییٹ کی خاط رکہراے دا نکی شب ریت حاصل ہو جا کی دواپچ او کا تفل اوردیع ا ہک کے جب جا 
کہ بیط ہرک دمیاادر جال وخوبصورقی ہےہاصل خوبصورتقی و جا تا خلا ق فا ضارکی خوصوری ے۔ 








فیوضات رضویه (جللٹم) جوْا_ ْ تشریحات عدايه 
اےمتلوم ودنا ےکر اگرالی نے اک رع کا شاد یضرف ا لے کک کرد دایئے دی اوراپنے چو کی انضلیت 
چاچتاہےاوددینکوتپد تا ہوقر ان تال اے ا یا ار ل ضرورعطاف اڑا کیک جوکو ین بھی او کے کی چک 
تر رتا ہت اڈ توالی اے ال سےبھی بہت عطافر اتا ہے "سو لکر یہی الہ بل >لم نے عدبیث میس ہمارگ راممأنی 
فربائی ہے :او رو لک مال علی لم انی خوائٹ سےکلا مو کرت ارک دی سے ذ با نکوفرکت دی ہیں- 
ال کتابیرے ا کا اباحت ٹل اہب ار ہر ۱ 
قال ابو بکر :اخصلف أھل العلم فیەء فروی عن الحسن ومجاھد وسعید بن عبد 
المزیز وابی بکر بن عبد الله بن أبی مریم کراہة ذلك ء وھو قول الٹوری .وقال 
أبو میسرۃ فی آخرین " :یجوز نکاجھا "ء 
. وھو قول أبی حنیفة وأبی یوسف ومحمد وزفر: .وروی عن أبی یوسف أنە کرهہ إذا 
کان مولاھا کافرا والدکاح جائز ؛ ویشبه أن یکون ذھب لی ان ولدھا یکون عبدا 
. لمولاھا وھو مسلم باسلام الاب ء کما یکرہ بیع العبد المسلم من الکافر ٠ ٠.‏ 
وقال مالك والأوزاعی والشافعی واللیث بن سعد *:لایجوز النکاح . ”والدلیل 
علی جوازہ جمیع ما ذکرنا من عموم الآیه فی الباب الذی قبلە الموجبة لجواز نکاح 
الأبة مسع وجود الطول إلی السحرۃ ء ودلالتھا علی جواز نکاح‌الأمة الکتابیة کھی 
علی إباجة نکاح المسلمة .ومما یختص مھا بالدلالة لی هذہ المسالة قوله عز 
وجل :( والمحصنات من الذین أوتوا الکتاب من قبلکم ) . 
جُزیعورت کے ساتھ کا کی ممانحتکا بین 
ولا وڑ تَزویخ الَْجييّتِ ِقزلہ صَلی الله علہ وَمَلَم نوا ِهم منةلفل 
الیكتاب قَیْرَ تَا کی یِسَالهم ولا کلی فَبَييِهِمْ ) 
خر ‫ٰ 
فورگزی عورت کےساتوشاو کرجا نی ہے ا کی ول می اکر لی ایی مکایقرمان ہے: ان کے ساتھائل 


‫ 


: 

















[ فیوضات رضویه (بلك) ۱ تشریحات مدايد -] 
کنا بکا اط رک ل رکھو الا نکیگودق کے راثیا شر داورا یذ نک ا 
علام۔ابن ہما مصتنی علیہ ال رح پت یں 
ملا نکا مکاح توسیہ بت برست ہآ فتاب برست ہتار: بس تکورت ےی ہوکنا خواہ یگ رت ل7ہ ہوں پایائیاں ٠‏ 
١‏ خز کا ساس یکافرہورت سے این ہوتا۔ (ناظری.٣ضش٣۳ءیررت)‏ 
جن ظا لد ہا احناف ے مال مکی ی لککھت ہیں - 
ملدمنۃ ٣ک‏ یں کسی ےکیں ہکا ء اگ مر ددکورت دوفوں ایک بی خرہب کے ہیں۔ )ود اورھراورے 
ملا نکامکاغ) یکنا ےگرچا ہی راس یں بہت ے مقاسدکادرواز ھتاہ گر جھا یوقت تک ےج ب کا 
ای ہب عبدد یت بانھراشمیت پرہوں اوراگرصرف نا مکی مودئی تھ رای ہول او رح نیرک اورد ج ری مب بھی ہیں کے 
1 مارکا کوئی رہب ہیس تن سے یا کیل ہوسکتاء نما نکاذ ہچ جائن گان کے بیہا لوڈ ہچ ەتا ابی ٠‏ 
کمابییے حا نکیا سے مگر جا جانے اورک شراب بزانے سے رسلا سے نے دارالھرب بی ا کر کے 
دارالاسلام می لا اذ ا باقی ر ہےگااورشود پآ یااسے وم ںجھوڑدیاتۃ میا و ٹگیا۔ 
(تارید کاب الفابٴء ح‌ال٢۶٥)‏ 
بتا مت یاصال فور ت کے تھا ۷اگ 
قَال ر وَا الْوَِيّاتِ) ِقَرلِ َال ر سر تہ 
تزْوِیغ الصَابنَاتِ ِنْ کانُواء نون بد 
(وَان گالُوا انز الْگُوَاِکب وَلا 
لاٹ وہ و کش یجاب لی تا مِْكاء 







فرمایازاور بہت برست ( ۶ورتان ہے سج ربھی شماد یکرنا چائز نیش ہے ا نکی دیحلی ال تھا یکا بیفرمانع ے: رق 
مش رک گودقں کے سات اح طہگ روج بکک دہ م وین نہ+وجا تل '۔صابیگدل کےس ا تحدشمادئیکرنا چئز ےکر یی ے " 
ری پرایمان رکھتے جہوں او رکا بکی حطاو تک تے ہوں' کین ا ضورت مل وہ ائ لکَا کا ححرغار ہوں میئیک ناگروہ 
ستابول کا اد تکراتے ہول اورال نک کوئی جرب کاب تق ان کے ساتوشاد اکنا ج میں ہوگا کیو د شر کشارہیں 
جے۔اس بارے میں جواختلا فمنقول ہے وہس صورت حال پل ہوگا جب اانکا ہب مشتبہ ذ2 راک نے ای کے مطای 





















جواب دا .جنر کاصودرتحال انا کے ما نے ٹوآ ادا یا زان کے ذ یج کےعلال ہونے اعم گا 


1 عووووؤ 


٤‏ 6 کو بے و دے۔ 

عم مؤیدة عبر من شر ولواٹمجیتکم و 
3 
و 








أريكَغز کی ار وَاللهُ بنفزارلی ْم ول اہ یه وَلَ ١‏ یه لاس 

َعَلَهْم ممَدَکْرزْہَ ۔(البقرء۱٢۲)‏ ۱ 

اورنٹرک وا یعورقوں ے اح رکرو ج بتک ملمان ن ہو“ میں اور یک سلرا نلوڈزیی مش کے انبھی اکر چو 
بھی ہدادزشرکوں کےا ند دوج بکک وواران ش لا ایک سلمان خلا مشررک ے اچھاے؟ اکر چرو ہیں ھتاہ 
دودوزغ کیاطرف بلاتت ہیں ۔اورالل جنت اورچشش کی رف بلاج کے اپ ےمم سے اورپ یآ حتٹ 


١‏ کرآئیں دوش حت ائیں۔ 


بت یسوی نشرلین ےنا عکاممانمتکایان ۔ 

صدرالا ال مولا ایم الین مرادآبادی علیہ الرم کھت ہیں _حخرت م مرن ایک بہادرٹ سید مال لی اللنعلی 
آلہ یلم نے یں مہ ممروانفر بای کرداں ےن ہی رکے ساتھسلمانو کال لاحیں دہاں عناقی نائی ایک ش رک یور تی 
جوزمانہ جاہلیت مج ان کے ساتحرحبت رکھ ھی ین اور ماللدایا جب ا کوا نکی کاخ ہوئی دہ پ کے پا آل ایر 
طااب وصال ہوئ یآ پ نے بخوف١الہی‏ اس سے اع را کیا اورفر ما کہ اسلام ا لکی انا یں دیتاحب اس نے نیا ں گی ٠‏ 


درخواس کی ؟ پ نےفربایاکہ گی رسول فد ال اللڈعلیہ دل یل مک اجاذت پرموقوف ہے اپ کام سے فاررأہو/جبآپ 


خرمیں ارس بیس حا ہوئۓ تو حا ل لن لک کے میا کا بات ددیاف تکاال پیآ یتنازل ہوئی۔(فقیراصل) 
اض علاء نے ف مایا کی فیک رم صلی اللغ علیہ لہ یلم کےس ات کڈرکرے ووشرک ہے خواو ان گو واج یکا ہواورۃ حدکا 


می ×(غازن) ۱ 
ایک رو زححفرتعبراللنہمن رواحہ نے سی خطاب ابق باندکی ککعما ادا پچ رخدمت ارس میس حاض رہوگ را سکاذکرکیاسید 


عال لی اللنعلی وآ زلم نے ا کا ال دد اخ تکیا عم کا کہ دواللغدکی دعدائیت او رتو کی رسال تک یگوائی دج ے۔ 


رمضان کے رفزےرعتی سےخوب دضسوکرلی ہےاورخماز یھت سےتضور نے فرمایادوعز مضہ ےآ پ نےعن کیا قد کانع جس 
نے1 پک انی بناکرمبحو تفر ماائی الکو ز اوک کے اس کے ساق ہا کرو لگا اور پ نے ایا کیا ال پرلوکوں نے طعتر 
نل لگ کیم نے ایک سیاہفام باندی کے ساتھ فا ا یں کن شارت تا لیے وا دی گے 















[ فیوضات رضویه (+لٹّ) ("4 [ 
مالدارشی ہے اس پنازل ہوا-۔ "َو شون می لان باندینش رک ےج ہے خواومش کی زادہواواین دا لکی وج 
سے !کی معلوم ہوتی ہو( ناشن الھ فان ءالبقر ۵ء۲۱٢‏ ۱ ۱ 

ران مرسی خی سک کور ت یش یھو رے پانھردیے نا ںکرکا ہے اما کے علا ہنی اوردین یلت رک وی 
عورت سے لان شا دینبی سکرسکتاا سکی دلیل الڈدتال یکا مند رج ذی ل فر مان ٰہے۔ ۹ 

سارک پ کیہ پچ بس تہارے لیے علا لکردئ گنی ہیں اورائ ی٣‏ نا بکاذپچتہارے لی عطال ہے اد ماراذ بچران 
کے لی علالی ہے اور پان سارانکوتی اور جو کت سے تاب دبے گے ہیں ا نکی ادا سنوی گن ال یں 
ج بک ان کےہپراداکر دا طر گرالن سے اتا عد ہیا کر دینش لکراطاضیز کر داپیشیدہبدکاری/د) (ا ر8( 6.) 

امام طبربی رای تھالی ال1 یت کتقی ری سک ہیں :( اورق سے پیچنہی کاب د گنی ےا نکا ادا نگو رش ) 
یی ا ےٹئ ٥لیا‏ علیہ یلم بایان لانے دا ےرب اود باقی سب لوزیٹ نیم تی لکتاب دکئی ہے ادردد رات اورتل پ 
تم لکرنے وانے بپھو دک اورعیسائی ہیں ا نکی زاداود یزامن گورتوں ےکی شا حکر سے ہو 

(جیمة یں ان کےہرااکردو) نی :جن مسلمان اورا نکتالی انام گورخوں ےت میا کر واو رئیش ان کے ہہر 
ادا دو(تفیر اطر ی( 6 0) 

اورمسلران مرد کے لیے سی وی میوٹء بت برست ٠‏ وخیمردکورت سے شا دیکرن علا یئ سکیوک ہاش تی نے کی ے 
مم مایاے۔ 

ا سکی یل مندرج ڈی لآ یت سے :الٹربماندوتا یکافر مان ہے:( اورقم مش رکیگورتوں سے اس وقتکک لکا نکر وجب 
ت کک ردوایران ٹیش لے تس +ا ود نلویڈیمش رکآ ذادگورت سے ب“بتر ہے اگ ہیں ایی گے ) اابقرہ( 221 ) ۔ 

مشرکعورت دو ہے جو بت پک رآ ہدج ہے دوعرب یل سے ہو اس اودقوم ے۔ 

اوسلمان عورت کے لی علال نی شک ووکسی خی سکم مرد سے شادی كرےء دہ شر یھو دی اورشہ ہی عیسائی اورنہ دی کی 
اورکاف سے شاو کی ے :زا ط رم من ئورت کے عطا فی کو وی کھودکی یھ ال ای اکیونسٹ اور بت برست 
وی ردے نیا حکرے, ال لکی ول التھا یکا فرمان ہے :( اویشرک مردوں کے کا می ای مود لکوت دہ ج بک کفکہدہ 
اییان نہ نے میں ءایمان دالا خلا مآ نشرک سے بت ہے ہویش رک یں اپچھاتی گے+ریلوگ کن مکی طرف بلاتے ہیں اورانڈر ۱ 
تذل امم سے جنت اوران یش کی طرف بلاتاہے+ووانیآ یا تلوکیں کے لیے مال فر مار اتا کرد شیحعت عاصل کر بی 
) بت8( 221 ) 

ما طبر رص الف رتوا لی ا سآ یت کی مس کیچ ہیں:( اوت مشرک مردوں کے نا می ارک کورق ںکونددوج بت ککہ 
دوایمان نہ لے میں ءاور مین غلامآ اشک سے ببتر ےگوہ ہیں اپچھاتی گے ) .فی تھا نے یہاں پر یمیا نکیاے 


۔7۔*ٗ۔“۔۔ں۔ں۔ں۔ں۔___ 





فیرضات رضویه (ملام) 27 تشریعات مدايه 
کہ :اتال نے مک نگودقول پیش رک مردوں ے پا کرنا تر کردا جا ہے د پیم رکا رک ہو اےموینو ابا 
موںکوان ک اش ضدو یتم ام ہے :اکا اڈ ن نام ےکرن جوا تال ادا کےرسول ماع دم 
اورنھا کی اش ریت پہایمان کت ہڑہارے یا اس سے ہت رہ ےکی ا نکافاں سی زاؤشٹرک مرد ےکر دا دہ نب 
ونب اوشرف والاي یو شہوواو یا کاشرف ای ا گے۔ 
دواد زم رکی کہم لی ےا ا کے اد شش ددایت جک :( اوقم ان وق کو یں کنا یں ددد) وہ 
کچ ٹیا :اپ دی دالے کے علاوو کی اوردین چا زویوری ہوا خیائی ادا رح مرک سے اپ وو کا ا کر 
ملا لیس ۔(تھی ار ی(2 ر 9ہو ) 


حا اما می انکر نے انیل 
ال خُر غرم وَلْخرتَا برح فی عالةلخراء4 رکال التَیٰ 
َحعکۂ ال بک جو وتزیخ زی لخرم ای علی ھا اللافِ لآ َرلُعَلی 
لعل رمک بل بی لغم رای 4را * رکم زی ٭ لی ال 
قلے سکم ََوع بَِيْزلَرَمْرَنخرۃ ۴(4 ' نا روا حول علی ری . 

تمہ 

فررپا: او حانت اترام وانے مرداورھالت اتمام دای کورت کے لے ہہ ات انس ےکردہعالت اترام می شاو یکر ٠‏ 

لی ۔ا ام شای علہال رہف رات ہیں:ییجائزٹش ہے ۔عالت انام والا وی اپ ولیک شاو کرک نے (یای سکرکا) 

ا نکی یی ابق اتلاف ہیام ش نی عل ار کی ریل نکی علیہ لمکا یفران ہے 'عالت اترام دش نہ 

اں کرےاور نکیا در ےکاکا کر وا مار دی دوروایت ہے: اکر لعل یلم نے جب سید و۷۸۷ 

ےتشر یکا آپ حالت ارام تے۔'دہوزدایت الا شیع لرعہ نے کیا ےا دہز کرنے گول 

٠ ہوگا۔‎ 


)١(‏ اخرج نسلم فی 'صحیحہ“٢/١٢٠٥۔۱۰۴۱‏ برقم )۱٤٤۹(‏ وابو داؤدفی ''ستنہ“ برقم )۱۸٤١(‏ والترمذی پرقم )۸٤۸(‏ والنسائی 





)۱٦٦١(‏ واین ماحہ فی ''سین“ برقم )١()۱۹۱١(‏ لیکماری فی 'صحیحہ“ ١١/6‏ برقم (۱۸۳۷) و مسلم فی صحیحہ“٢/١٢۱۰‏ برقم 
)۱٣٤١(‏ وابو داژد برقم() ۱۸٤‏ ولٹرمذی برقم( )۸٥‏ والنسائی فی ''المحنی“ برقم (۱۸۲) واین ماحہ برقم )۱۹۹١(‏ 


عالت اترام کنیا میں راہب اریہ 
جعفرتعثان شیا رعھ راو 4 کر دسو یکم لی اٹ علی دا لم نےفرنیاکہی ماس ب یل سح کی ما اگرے 


[ فیرضات رضویه (بلم) 
اط رت(دلاییاءکال:) تھے غورف زجلددوم: حدی لم 12928 12 

حطرت امام شاف اوران خلا ء کے ززد یک خودانا یا کر نے یاس یکا ا حکرال ےکی ممانخت کرد یا کےاخود پر ہاور 
یی مرن ےک یمالنخت مرو دج یی کےعور ہ ہے۔ تا خرن ھخراتف نزو کات اما شش جا خداچا نا حکرناورست 
اور دہ یکا فا ں۸ناجائڑے- 

ر اہی مرا مکی وا ضف با نے ما ام ایا 
درستتہوگا۔ 

حخرت ام ئعمبوعیزہکے اں تیو ںک مازمتصرفکرددت یی سطود پر ہے ءا نک یل یی ےک حضرینلل بط 
علیہ دا لہ یلم نے اترا مکی حالت ین تعفرت لیو نہ شی انڈرکٹپاے اپنا کا عکیا تھا 


(زاہب اربب ۳ ل۳۴ ادقاف مخاب) 








حالت اترام کے ناب می ف نٹ یکا گکایان 
حضرت ان عباس شی ایر کے ہی کن یکر سی ال علیہ دا ہویم نے تحفرت ون شی الڈرختہاسے اس حالت مل 
نیا حکیاکیآپ(عمرۃ القضا کا ) ارام باند تھ ہوۓ تھے ۔(بفاری سکم ہکوہ شریف: جلرددم : حدی ٹہ ۱۹۴۹) 
حرت یز یدین ام (نا لی ) جوا ما وم نت نیمونہ یی الکن پاکے بھاقئج ہیں اتی خالہ رت میموں شی الکتہا 
یق کرت ہی ںک سو لکری می ا علیہ د لہ کم نے ان( ہت ممون ری اشکنہا) سے جب نا عکیا لآ پںی ال 
علیۃآلہ یلم اترا مکی حالت ریس تھے ۔(محکووشریف:جلددوم:حدیٹلہر 1230 1+م) 
حفرت اما گی لن رح ال عیفر بات ہی ںک ک لا زی حصفرت ایا نشم اوعیفہکےعلادہ) اس بات کنل یں 
حضرت لی الیل علید لہ یلم نے جب رت یھو شی لطعت باے نا حعکیاق ال وق ت7 پیل ا شعلیہدآ روم واات 
اترام نیس تھے.ہاں حضرت لیو شی ای رعنہا کے اتآ پ مکی علیہ د لہا کم کنیا کاانخہارعا ماس وت بواجب 
پم٥لی‏ الف علیہ وآلہ زلم اتراممکی حالف یل تہ پا رآ پ اشن زلم نے فحفرت میو نشی ال رعتہا کے ساخوشب 
زفاف مقام رف دی یش جک کےراستریش داع اس وق تگز ار ج بک پم٥لی‏ انعلی دہ نیلم اتا کنل چے ج_ 
نیبعدیٹ جسےجرزت میوتہ شی اٹمن کے بچھا تج ععظرت یزیر نے رای تکیا ہے :نت ان عبائس زشی ارح ہی ال 
ردایت کے پاٹل برخلاف ہے جوا سے پا لک یی رنعفیت این ع اس ڈشی ال کی روا یت لس یا تکوغاب ت کل ےک 
1 تحضر تی اولرعلی ہآ ای نے ححفر ت میمونہ ری وڈ نہ سے عامت ۱71م میس ما کیا اج بکہطرت بز یک برروامت 
ال پردلالتکرثی ےک تعفر تی ون شی انا ےآ پ مکی علیہ دآلردسل مک ا ال وت ہواتھاج بک یآ پصل اف علیر 
و لہ یکم حالت اترام فیس تھے۔ اط رح ان دوٰوں روایقول شی تال ہوگیاے- 





. 'صسسس۱تککصعع سےچ جج <کپ و ے.ووچکتیت_یکع۰-۔وو۔-ت---9وہت- آ 
تورواوت 7 









[ فیوضات رضویه (ملںم) ۳۳۰۳ی : تشریحات ھدايه ۹ 
نیرت ان نائ ال شی ارح کی روا تکوتر دی ہیں او ل زا وج ےکہتعرت این انس دش اریت ام 
فشل رقوت حعافظہ فی یرت اوراپٹی شالن مرتبت کے اتتبار سےجضرت ید پیل زیادہب گا حاصئل ہے دوصسرے کہ 
حضرت امی نک با ال شیا ال نکی روای تکوہاری سکم دفو نے لکاے ج بک حضرت :یدک روا تکاصرف سے ضٍ 
کیاے۔ 
۱ اب رای ہی با تاقلفرت نان نافع ردایت(پار) اما مکی حالت یں نیا کر ےکران ےکی ممانعتہۂہنقول 
ہے؟ قرای کے بارے می نیعلا کھت ہی کہا لعمافعت سے بیمراد یی ہےک زی نکر اکراا ان ایا ترام ہے۔ لہ 
ا کا ظا ہرکرناہےکیگرم چوک ہا کعبارت می ول جا ہےاس لئ ا کی شان اوراس کے عال کے اسب کیل 
ہ ےک دہ نا حککرے پا اکا کا کراے۔ چناج راس دی کشر می دضاح تک کہ یہاں ا لعمانع تکا 
مطلپکر زی ے۔ ‏ ۱ : ۱ 
جخرت۴امامگی النۃکے بالفاظ وظھسر اسر تسزوسجھا وہو محرم (جحضرتئیہوتہ شی الین اک اج پ کے 
شیا کا ظہارعا ماس دنت ہواج بک یآ پیل ال علیہ دآلہدیلم اترام کی حالت یش تے۔ -- 
دراسل شوانع کی طرف سےححضرت ان عباس شی یشرع ہکی اس دروای تک ۔آ پ مکی علیہ لہ وملم نے تحفرت نیموتہ 
: شی الشرعن سے اس حالت می میا حکیاک ہآ پملی ال علیہ لہ یل اترام باند ھے ہوئۓ تھے ۔کی تاد یی ہ ےکآ حضرت یی 
الہ ال یکم نے کیا تاس وقت کیا تاج بک یآ پل الف حلی لہ لم حالت اترام رڈنا تے ہاں اس لیا کل( 
لوگ ںکواس وقت ہواجج بآ پیل ال علیہ ول ہویم نے اترام با ند حلیاتھال 
اما گی انت ظا ہرک را ات یل رنفرت این عپاں رنھی ال یھی اس مکاح پا علم اس وقت ہواج بک آ پل الد 
علی یلم والت ارام یش تھےاس لئے دو بی یجےک یا آ پل لی لہ لم نے حالت ارام جی یکاہ حالاکلہ 
شوان کی طرف ےححفرت ان عامس زی یدک ردای تک ہیتا دی لف سے زیادوکی حیقی تی ری 
ححفرت ابواج شی ابشرع کے ہی ںکرسو لک رسکی ال عل یل یلم نے جب ححطرت ون رش الڈدعتہا سےا ںکیاھ 
آ پملی ال علیہ لہ لم حاات اترام نویس تھے اورجب التا کےساتوشب زفا گزادیی تب بھی حالت اترام می یل 
تے۔ نان دونوں کے درمیان ذیاع کا نام نے چانے والا جس تھا۔(ا ہہت خ رکیپ امت نرک نے فرایاس ےکر بیحدی ث کنا 
ے۔( موچ شریف:جلردوم:حد یٹم 1242) 
حدیر بھی عظر رت ابن عپاس شی الیل رع ہی ال ددایت کے برخلاف ہ ےئ میس ععقول ہے تحضرتت لی علیہ 
یلم نے حر تمیوز شی ڈرخناسے ڈیئاس وت کیاقا جب کآپ“ لی اش علی ول یلم حالت اترام یل تھے ءا 
٠‏ مو برکھی یجان می ےک یتر ت ان ع راس زی الع کی ردای تکو فا اورسلم نے لکیاہے جب راس روا تکوان دیون 













فیں ضات رضویه (لنم) (4۲ 
وی سے بیعش 
لئ تع ححفرت ای عراس شی الڈرعف کی روا تکوحاصل ہوگا- 
ج بن ارسی یکین سے ہوقاعدوفقبیر ْ: 
ج یک اٹ زاس سے ہو جےآحی دن سے پان جاے ایز ے ہو کاحال مت ہکن یلوم ہوک راوی 
نے ول مھرفت پرا کیا الف ی انبا تکرح ہوگی دی .( انی ) 
ا سکاشوت بے سے حخفر رت ان بن عفان شی ال عنہ بیائ نکر تے خی ں٣‏ کب سول ائظر یھ نے ف ایا 2 اجنانکا ںکرکا 
ہے نی اکا فا کا ینا مد کے ۔(مسلم ا۴۵۳ بب نا کاگا)_۔ 
ای حہ بیث میس ہہ بیا نک امیا ےک حالت ا ام یل کان کیا جائے از یہاںامکائی مان ہد ےج کا دس رک رٹل 
سے عال مضتہ لہ ایی اشجا تک رح ہوگیاوردودوس ری ردایت ہرےے۔ 
ححضت بن عپائس رش الاجا گر تے ہیں" کررسول اللد نے حال تا اترام ٹس" ہریت میمون زی اش کہا 
سےا عکیا۔( یلم۵۳۱ ظز اکب اض ایل ) 
اس رایت سے ہنی دالی ردای تک عا لمشتی چیہ ایک تس رک ردایت ٹل ہے چھ بن یجن اکم وا نکرتے ہی ںکنتقرت 
میون یی اوڈرعتہانے بج سے یا نکیا کررسول اوڈز خنے بد تے ال ہون کی عالت یش شا کیا بلفرت لیو یرگ 
ورای اس زشی ایڈیٹی: مکی ناییں .لس لمجا ہکتاب النگا قرب کب خا کرات ) 
ملمان با٣‏ لکتاب باندیی سے نیا کر ن کابیالن 
جویمززْتزریع ااموفنیعة نٹ آز کیک َال شی رَحمَة الله لا جو 
۲ 9 جار نگاجع َمَاء صَرُورِیٔ عِنكهلِمَا یه مِنْتَمِیضِ 
الْجَْزء عَلی الرٍقِ ء وڈ الع الضْرُورَةبالْمسْلمَةوَِھَا جَعَل طول الْكرَوِمَایمَ 
ره رك نل یع الَصْل فََکُزْن کہ الا يْعَضِل ارس . 





یی 


جم ٌ 

نی رکے ات شاد قکرن ا ئز ہے خواودومسطران ہو کی ہوسا مم شاف فراتے میں :آ زائی کے لے ہہ بات چائز 
ٹیس جےکددہ کیٹ کنا بیگورت کے مات شاد یکر ے۔ائ کی وج یہ ہے :النا کے ند ی ککنیٹرکے ساتخ ناکرا ضرورت 
کے وقت جائز ہوتا ہے یگ اس صورت میس آ7 زاوکو ای بی لکزنالاذمآ جاہےاو سک کورت کے ذ ری یضر وررت نم مکی : 




















فیوضات رضویه (جلٹم) تشریحات هدايه ٠‏ 
ہے۔ ا لک وج اگ ہے آ زا ددرت کے ساوشاد کر ےک استطاعت رگاس کے لے رکاوٹ بڑگ۔ مارگ لی ہی 
ہو مطلق ہے کی سک تی مفلق سےاوراس میں7 زاوج کےتسول سے ردکتالاف مآ را کے اےخلام منانالاز مآ 
اذ اجب ووامص٥‏ لکوعا اس کر قودص کی حا اص٥‏ لکرے دالاتہوگا- 
پا ندیکوآز اک کے نیا حکرن ےکی فضیلتکا یالن 

حفرت ابوبردو شی الڈرننے اپ باپ کے والے کیا سول اڈیلی ا علہ لم نے فا اکیت یچس میں شن 
کے نے ددکنااتھ ہے۔ ایک دہ جا لکناب سے ہواورانپنے خی پر اور ٥ل‏ الشعلیہ کیم بایان لا اور( دوسرے) دہخلا مج 
پآ ا اودالش( دذوں) کات اداکرےاو( قیہرے) دو یجس کے پا کوک لیر +و۔ جس سے شب پا یکرتاہے 
اوراےتر بت دےاذاٹھی تر بیت رے پیم رےذ لیم دنےبچھراسےآ اوک کے اس سے نا اکر ئےہو اس کے لیے دو 
گناہ ہے گل رعامرنے( صائؾ یا سے ) کیاکرہ نے بعد نٹتھیں پیراجرت کے ادگ ےل ودض) ال ے۴ 
حدیث کے لی میک ککاسفرکیاجاتاتھاد : 
حدبیٹ ے ہا بک عطاقت کے لے لو یکا ذکرص رع موجود سے اؤ بیو یکوائی پ ریا لکیاگیا ہے۔ ان لکاب سے بد 
سا یی مراد میں جخضوں نے الام قو لکیا۔ اس حدیث سے بھی معلوم ہوڈمنیم کے اترتا یب تق اد بکھااادرگدہ 
۱ تزبیتدد ینائگی ضروریے۔ _ : 
ند کے ئا کے بح دآزادسے کا کمن ۱ 
عل جا ال بای علہار مھ ہیں ۔ پل با نی ے یا کیا پک رآ اق دفوں پیا ہے ورگ ا نکی سے پا 
اجاز تم الکؤب کیا اوردخول شرکیاتھا بآ ذاشدرت* سے نیا ںیا اب ای کے ا الک نےاجازتدگل67ا تہ وا لی 
اگرفلام نے پقیراجازت مو7 دےفار کیااوروخو لکیا نچ ہا ند س ےئا عکیاءابب موی نے دوٹوں نا گی اجازت دک 
٢‏ دی ناب تا زادکور تکوطاا قی دے دک یتو جب کک دوعد ت نل ےہا نی ےنا ہی ںک رسک اکر چ ین طلا قیں 
درے ری ہلان ۱ 
ارت :اح یس زرہ+وق نی ے ایاج چائز سے اکر چرالی استطاعت ہ ےکآ ذادکورت سے ار کر نے باند فا 
میتی اےطلاق رج د ےکآ زار ے کا حکیاء گر رجح تک ٹالدہیا نری رز یی گر ولوپ آناہ 
عودٹقں ایک عق می ایا عکیاتذ بن یو ںکا+وگیااددآ زاگورلز ںکادہوااوروڈل چارچارگ لآ ژاوگورلڑ ںکاہواءپار لو لکا 
مسیومتکبفض) -- ٌ 
ٰ زومرں ے٣”ق|جَا‏ فا 












فیرضات رضویه (لثم) (4۳۱ 
وَایکغوا اتی نک َالش لتق ین تدم وَالِکم إن کک وثوالقَزَاء ہمان تَطلد َال 
وَاىعٌ عَليمٌ ۔(النور ۳۲۰) 6 ۱ 
اوداِپیقو مکی بی وئوقں کےا حکردیاکرواواپنے فلاموں اورونڈریوں کےبھی جوئیک ہوں ( ا مک دیاکرد) کرو 
ملس ہوں ےق زداا نکوا نل ے خشوا لکردےگااورشدالء ہت ) وسعت دالا اد( سب ھم جائے دالا سے 
.اس نی اتی نے بہت سے اکا مان ماد ہے میں اولا یا کا علاءکی ماع تکا ضا کہ جیأل نا نکی 
قزر ت رکتا ہواس پرنیا ںکرناواجب سے تضوسلی ایل لی یل مکاارشاد ہ ےک را ےو جواپو ات یں ے جس نیا اکاطاتت 
رکمتاہوءاے یا حکر دنا چا یئ _ مکاح نرک تی رک والاش رگا کو چانے والا ہے اور جشے طات نہ ہددہ لا زی وذ پرروزے 
.ٹیا کے لیڈٹی ہد ری مسم) - 
ملین می ہآ پفرماتے ہیں زیادواولاشن سے ہو ےکی اید ہوان سے یا گر اکنل بڑ ھے می تمہارے سات اور 
او م ٹف رکر نے ول ہوں ۔ ایک روایف ینم ہے یہاںن کفکہ چےکرے ہوے ہ چک کے سا گیا یی ای مکی 
ج ہی کی ہیں ایل لت کے نزد یک بیو یکامرداو را رخماوند یئور تک "ام کھچے ہیں ہخوا٤ددشادی‏ شدوہویاغیم 
شادکی شدہ ہو ۔ بل رمیدرقبت دلا تے ہو راتا ےکر گر کی نبھی ہوں کےتذ الکن انل وکرم سے امدار بنازے 
گا خواود ہآ زادہوں خوا:فلام ہوں صد بی کب ریش الشرح نک قول تم اع کے بارے یں الل کا عم مادءد وم ے اپنادعدہپورا 
مر ےگا این سحوددضی اق خنفر مات ہیں امیر یکوئا میں طل بکر. رسول انڈیسلی ای عیفر ماتے ہیں :جیاتم 
کلوکو کیا مددکالل کے ےن ہے۔ ا حہکرنے دالا جوقرا مار سے نی ھکیکمیت سے کا حکرے۔ دوکصتت اکھد د ہے والا 
امت کاارادوادا شن یکا ہد دوغیازیی جو ال کی رو یش ملا لت مرگ وقیر) ٠‏ 
اک ت دی دوردایت ہے جس بیس ہ کول انڈی اٹ علیہ یلم نے ا ہش کا نا ای ککورت سےگرادیانٹںس 
کے پا وا ےد کے اود یھن ا یہا ںت ککرل دہ ےکی نگ بھی اس کے پا ےی ٹک یھی ا فق ری او سی کے پاوجود 
آپنے ال کا ئا حکردیااددھ یراک ہجوت رآن اسے یادہے ٣ای‏ وکا یادکرادے۔میای ہا کرناری الل سففل وکرم 
پچ ںکوما الک ایس وسعت د ےگا اوران روزی پان اکا سے اورا کی بیو یکوذالت 6۔ایک حد یٹ اکٹ لوگ وار وکیا 
کرت ہی ںکرفقی ری می بھی یا حکیاکروانڈش می کرد ےگا ۱ 
عافطائ نیک رھ ہیں ۔ مر ڈگاو سو بعد یٹ لگز ری نی وی سد سے نشیف سندے ۔اورن گیل ال لاپ 
روابیت کےا لمشیمونن می لکوئی ضردرت ہ کون ت رآ نکی ا لآ یتبادران احادیٹ یل بی چزموجودے- 
رگم دیاک یچ نہیں خحاح کامقنروزنیس دوترا مکاری سےکیڑیں حخورلی انڈرعلیہ یف مات ہیں اے جوان لوگ تم میں 
سے جونکا کی دسمت رکتے ہو : وا حکرلیش ہیڈگا ہگ یکرنے والا مگ کو پچانے والا ہے اور جے ا لک طاقت تد ہوو و 


نز نے ول 












و ضات١ط‏ 3 
[ فیں ات رضویه (برمم) 
پے زےدوذوںکارکنا رود کر لے بی اس کے ل تھی ہوناہے۔ یی ےج یت ال س خائل 


ےتا یفرمانآ عت(وسن یستطع مفکم طو لام یں لویڈریوں ےاجاعکرنے سےم کر پہترہے۔اس ےکسا 
صورت من اولاد پر ملا یکا7ر فآ جا ہے ۔( تق ای نکش الو"س) 
ہوگیادہا دک کے ست ران کابیان ۱ 

رت رین اگیم اذ وللدتخزتتگم سے اور وہب کے دادا رت محاوب باب جید) سے رداع تکرتے ژ کہ 
سو لکری می ال علیہ لم نے فربا ےکی چامترچھپاے رکوعلا دای یوک بای اون کے( کان کے ساٹ اپناست چنا 
نردریکئیل ہے) رت ماد یکچ ہیکرش نے کیاکہ باسول لیدع ہل اھ جا ےکآ یی جس ناوت 
تھائی می ہو کیاد ا چیا اپناست چھپائے رکے؟ 7 پملی علیہ لم نے ربیل تھالی لان تر ہیاس ےش مک جائۓے 
(ت فی ءابوداوداین اج مو وشریف :جارس م:حد یٹم 336) 

پیل ال علیہ یلم کے جوا بکا مطلب ہہ سےکرخلوت می اکر پکوئی موجوڈیس ہونایان اسوق تکھی انا کنا 
مناسب یل ہ ےکیونلین تال ہہرصورت د تاس جھاضاوں ز دا بات الکن ای ےش ھا ایا جائےہذا 
اس سے لوس ہوا اکخلوت مں/ ھی مرکو جم چھپاے رکا داجب ہے ہا سض در تک ہنا پرکھولنا چان ہے۔ 

حدیث ت یں سترکو چھپانے کا ام دراگیا ہے اراس سمل ہم وی آورلونڑ یکا چواسشنا وکیا کیا ے سک كی یدگ یااپالیڈل 
کے سامئے اپاستز چنا ضردرئی ننس ہراس سے ہ بات داما و کرلک ادا چان شی مردزشورت کے لے اک 
دسرے کست رک طرف نکیا غاکردپےئیں۔ 


آزاد وٹ کے ہوتے ہو ےکنیٹرسے ئا کا ۱ 
(رلَیترَرَجْاََةً علی حْرق) قزل صَلَی الله عَليِ ولغ ات طلی' 
سیت " وَهُو مُرَبِطْلاقو حُجَة لی القّاؤي رَحمَة الله ِیتَجريزو ذِِكَ 
لئے مَإلِلٍِ فی تجُوَیزِہ ذِلِكَ برِصَّا الْعْرٰة تلق را فِیْ 
تَنْمِیْف انی لنچزن ہاب و کھظئک طز 
الَحَیْافیٰ حَالة الِْرَ ادِفُرْ حَالے انظِمَم رم اعرجدلدر نی اص ۴۱ل لاق 


جھمم 
ھرپأ زادید کیم وجودگی می کی کے ات شاو سکر ےگا کی مل بکرم لعل لمکا فرمان ہے“ زاد 

















[ٍ فیوضات رضویه ميغكم) تشریحات مدايه ( 
بیو یک موجدگی مکی ر کے اتھشاوی دک جائے'۔یفرما: اپ اطلاقی کے اقبار سے اما شی کے خلاف جت ہے کل 
دوفلام کے لئ اس با تکو جائزقراردہیے طیں۔اود ماما ک تفلا ف بھی جت ے کیونکدو ہ1 اد پیوئ کا رض منری کے 
ساتداسے جائقرادہتے ہیں ۔ائ کی ایک ول بیھی ہے :ا ک ایک دہ یہ ہے :ظلا ید تکونصفکر نے ہی اث انداز ہو 
کے جی اک ”تاب اعلاق ہش اس پنر ہیں بشکریں گے زا سکی و سے انرائی حالبت م۲ لکی علت ثابت ہ 
جا ۓےگی نکی ا خلا مکی حالت یش ہوگی- : 
خلا قو نکیحعصست می موشنیں چی یقرت می مور ہولی ہے۔(الحسائی) 
فتپائے احاف کےنز دک بجی اعد کشر نے خلا لکردیاقلام کے تما ا آ ذو لکردیا ےگا 
کیو نکوفمت می ‌اٹسی مساوات ہی جس می خلامیتکاکوئی انی ا داش مرخ آزاٹس کےقصائ ہے ای طرح ٠‏ 
لام کے ون بی تما بوگا جلاک یکا ثرد یتم اش ردروتاسےک خلا گی دیت ول دداہ گیا ںکاشوت ہے 
: ترجمہ:او را مل آتہارے لے زنی ے-(الیقرہ )٢١۹:‏ 
.ا سآیت م موئ یگ میا نکیاگیا ےج یش پرآزاددظام بزمردوورت سب داش ہیں۔ حضریتگی او تفر ت این سحودرشی ٠‏ 
این مانےف ایا ہ ےک جب کو یآ ایفام کرد ےتال نے تسا لیاجا ۓگا نف بن اب یشیب ج۳۰۶ ادرۃ ارآ نکای) 
خلامی تک ا ھآفریی: 
خلائی ایک ایی اش رآ فرریں حالت ہے ج سکی وعسے انسانی وق می در ےتبدل فی رونا ے۔ 
چا درف ریی ضر ء ما لمت سے عطہ دنر دوتماماحوال می کہ چہال غلام کے توق اورآ راد ےق کے درمیان و" 2 
فر قفظ رآ جا ہے پگ شادی میا کے جونطرقیتقاتے ہیں دہ بھی حالت خلامیت یش بہت سے تخزق جآزادلوکوں یف ہیں 
فلاموں کےا قداوا لکی وج سے اسلام نے ای ںآ ری دیاش آ راوگ دای ےکم دی ددصرےآزادانانو ںی طز 
اپ نگ ضسرکریی۔ 
تا خی ر146 
وا نقطعت ا ولایات کلھا بالرق ء(الحسامی ) 
لام تک وج ےقام ولایاتثخ ہوجال ؤں- 
رم کےمطابق فلا انتا نات سے عاجز ہنا ےکک دہ یگ شی اپ ا الک ک ےگ کے اف رونا اورجپ 
اسے اپ اویرولا یت ھاصک یل ہا دروسروں بی ولایت عا مل نہہوگی اس لن ےک اد کی دا مت سب سے پل خو دا کی 


ے......۔..۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔.۔۔_۱ '؛۱٣٣'٠[ت”-ک_‌کسےععیے-سے۔۔ےسھت*ے-*۔-.۔9.۔-۔--.ح‏ دویوےےے۔۔ [۔۔۔ 











9٦ 


۱ 
ے ح 
ات رایت ہوکی ہے گردوروں ایت ہوقی ہے۔ " 2 
اکا ٹم وت ہہ ہے جعفر تعد اق نگرریتی الع نیا نکرتے خی ںکحترت حا کصدی نی اڈ عتاانے ارادوف لیا 
کیک با کو زا کردوں ‏ چک می کے انکوں کیک ہہمپ وا شیا رق روش تکر سی گٴٴ رایادل مادے 
لئے ہوگی ل(حخرت ھائش تی ان ڈیکتھاف بات ہیں نے ا کارسول و میٹ سے ذکرکیا۔آپ نے فر ایام ا لکوفقریدنے 
سےمتر ولا رفآ ذاوکرنے دا اح ہے( صسلم ا ص۹۳ ء2 کب نا زی ) 
آزادد پان یکواب می ش رن یکاہ تکایان ۱ 


حر ت ہار بن ع با او رکبد شی عم سےسوال ہواکہای کٹ کے جیا می ل7 زاوکورت موجود ہو مرو وکونڈی ے 


ا کناچا جواب دیاان دوفو ل لجع کرد ہے ۔(خوطاامام اک: ططراول:حدیٹیم 1004) 
جحفرت یمن سیق ب مت ےکآ زادثورت کے ہدتے ہو قے لوط کے تام درکیا جا ےگانگرجبآ ترازقورت رای 
: ہوا دددان ناوراک کے پا رہ ےگا اورایک دن لوٹ کے پال- 
ححضرت ما الک نے فریا:1 ترادگورت سے اکا حکرن ےکی ذد رت ہو لویڑ اکا ضکرے اوراگ ر1 زاق٦ارت‏ ےکا 


نے کی فررت تو تھی لوک سے اکا نکر ےگ راس حائل می سک ڑنا کا خرف ہوکینک ال جلاارنے فرایاک جنت ‌ 
یس سےففررت تر ےک زالاںکرآل ےاج رن کی ملما نمور وں ے نیا ح کر نےاورییا' اں ٹس کے واسلے سے 


جقم یش سے نا کاخو فکرے۔(عوطاما مالک :جلداول:حد یٹم 1005) 


علا .ملا ولب نکی عل ال رح بگگت ؤں_ 
آ زادگورت ثحائ می ہے اود باندکی سے ا کیا نہہوا۔ لی ایک مقرمس ددنول ے با کیا تہ رک ا جوا یاھری 
ےشاروا۔د 


ایک عمقدی آ زادورت اور با نکی سے یا عکیااودی وج ےآ زادگرتکا ا نہ ہوات ا عرگی سے نام ہو جاۓے 

گا۔ پیل با کی سے نیا نکیا پگ رآ زاد سے دوفوں ما ہو یئاوراک دی سے جلا ات مالک یا حکیااردخوی تکیاتھ پر 

آزادفورت سے کا حکیاء اب ال کے ما لک نے اجازت دن فا نہھا۔ ی1ک رفلامنے برا پازت مو7 ء ےکا 

کیااوردخو لکیا پچ ربا ند ے نا حکیاءاب ول ے دوول ا ںک اجا تک ۃبای ےا ہوا- آزارکور تلطلاق 

٠‏ دے دیی اف ج بکگک ددع ت مل ہے پا گے نیا ن۰ی سکرکا اک ین طلا یں دے دی ہوں۔ اگ ر7 لاح میں ن ہوتو 
ا نیا ےا از سے اکر اتی اتتطاعت ہس ےکآ ذاوورت سے گا کرنے۔ 

ادداگرہا نری میا ھی ا سے طلاقی رت اد ےکآ زادے ڈیا کیا رجح تک تو دوب حری بدستورزوجہہوگئی ۔اگر پار 

پا ول اور یا ا زادگورتں ے ایک عق موا ںکیاپا نو لکاہوگیااورآزارورل لکا:بوااوردووں پارچاڑشش17 زار 


ہی ۔‌ٰ‌ ىثے: 2 


ہمے‌٥‏ .ےت 






فیوضات رضویه (+امث) ٠‏ 
حور ںگاہواءپا مو ںکانہوا۔(درختا ہکا ب انا ۷ )٤۳۵۰۶۷٢۴/٢‏ 
آزاددا ند یکوگ کرنے م فی خراہبکامیان 
دا شایانے یہ بات یا نکی نے شور ذارد ودای رکا لین کرو نو سے 
عورت ہدک ہو کی موجووگی می مس یکن کے ساتھبھی شاد یکر سکناے۔ 
امام شاف یی کادیل ےآ زاومرد کے سے ش7 7ز و کی موجودگی م شس یکنفر کے ات نیا کمن ےکا 
. عمانشت شو ہرک وجہ سے ہے لی اکرش ہآ زاد ہگ کنیٹ رکے ساتھ نیا حکرنے کی صورت مھ دص ان اولا تاوفلام 
بنانے والا ہوگا“' آیبرستں ے۔ 
رن جب شوپ روددی فلا وا تق اب ای صودرت یس ہہ جال شاء زس ہوگی اس لئے ای خلا می1 نادیرل 
موجود وو کیٹ ےہا اتدشاد یک رکاے۔ 
تماما الک ا بات کے ئل ہیں ۔ ارآ زاوثورت نیک ال با تکااعانت دےد بچ ہے فیا درس تل مکیا 
جآ ۓگا۔نواہشو ہرآ زا نی ہو اسیک لام ہا نکایکہناے: 1 زازکورت بیو لک مو جووگی می کنیٹ رگ ساتھشاد یک 
مان تک ربعرف٦ٴ‏ زا وو کات بے جب دوخوداچاج ساقذکرنے کے لے تا ہے را کی ما تک وج 
پاٹ یں رگی۔ 
اتاف نے یہبات جیا نکیا ہے۔ نی رپ نے لی طور برا رشارفرایاے۔' “زا ور تکی مو جودگی می س کی ر ' 
کے ساتحزلکاب نکیا جائے“۔_ 
اج دا تح شود یراس با تک مافحت کی کہ پیل ےآ زازکورت بیوگی موجودہ نت طکنی کے ات فا ں نہیں 
کیا چامکنا۔ اس حدیت میں شوہ رکے فلام ہونے یآ زاد ہو نے ا آ زادگورت بیدئ کیا ریضامندریأ یا عم رض مندگی کے 
حوالے ےکوی شرط ان کان ٛے- 
اس کے بعد مصنف نے ا لک دوس ری و رش ہے میا نکیا ے: لام ہونے کے نیج می امت نصف ہوعالی ے۔ 
تی ےآ زادمرد بیک وقت چا رخواتن کے سا تنک حکرسکتاے لین فلام کے لیلحت نصف ہوجالی ےاورووصرف وو 
زا ئکرسکنا انت یا توانے اہر مو یضرف فراری جات ںی جب کن بھی شاو کرنے 
لا تد ہنی کے اتا حکرسکتا ےلیک ن انا مکی صورت میں شی پپلے ےآ زاکورت بیگ مو جوشی دنس کے 
ساتحدد دی ویش لکن ےکصورت ماس کے نکی کے اتوید یکرن نہیں ہگا۔ 
ایا بارعا مرن فکگ اکا سے اس کے خلا فآ زازثورت کےساتھانفرادی عالت مل شاد ک چا 
0-0-7 ے تھے 












[ فیوضات رضوید (لكث) 
تی ےاورانغا مکی حالت می بھی شا کی اق ہے۔ 
کروی یا موھد می سآ زراذگورت سے اکا کا 1 
(رتَجْزْزتَرْرخ مرو علریہ يَقَرُبے صلی الله علي زلم <وَتكخ الخرَةُعلی 
ات سے مک او وا لع 
ات4(١)‏ " تھا ین النْعللاتِ فی نع العالاتِ لا تقد فی عَقَِا ۔ 
> من : ١‏ 2 
اود باند یک موجوول ٹس زادفورت کے ساتجھ شاو یکرنا جائتز ہے ا کی ویل می اکر ضلی الل علیہ ییل کا یف رین 
ہے کیٹ ( وی )کیم جو دی مٹ آ زادکورت کے ساتھ ا عکیاچاسکن ہے''۔ا لک وجہ بای ہے :دہ ہطر ع کی عالت من 
علالی ہے اودراسں ک ےت کوخص فکرنے وا یکوئی وی ہے_ 


)١(‏ اخترجه الدار قطنی فی ”سنہ“ ٤٤ء‏ عن عائشة رضی الله عتھا بسند ضعیف' وعند'الطبری عن الحسن مرسلا: "ان البی ثّ قال: 


۔. ”وپنکح الحرۃ علی الامۃ" موقوفا علی جاہر بسند صحیح انظر'"نصب الرایة“ ۱۷٢/۴‏ و "اقدرایة“ ٠۷/٦‏ 


آزاوقورت سے کا کن ےکی امیت 


کٌ جحفرت ا سککتے ہی ںکرسو کری سی لعل یلم نے ف ایا جیٹس اس با تکاوا+ضنرہ+وگ۔:+ز:ا نباصت ے پاگا ۱ 


کی حات می اور ایز ہانڈتھالی سے ملاقا تکر ےھ اسے چا ہی ےکآ زا وق ےہک حںکرے- . 
(مگوہشریفف: حلسم :حدی ٹنم ۲06( 
ا سک وجرعا لور رآ زاوکو رٹ شلوڈیو کی ہت زیادہ پک وہای ہوفی ہیں ال ا نکی کی کی خالطت دمباشرت 
کے ذدییرا نکی شو ہروں مس سای تکر نی ہے پھر یک ہآ اور اپ اولا وو جوادب وسلیقراورتہف یب اتی ہی وولونڑییں 
کے کی باتأئیس ہ ےکرونکہ جب دو شودکھ کت ولیست حیثیت ہولی می تو ای اولا وکوادرب وتہذ یب اوراخلاقی ‏ ےکس ےم بی کر 
٦ 239000‏ 
حضتگرہ وب شعیب اپن دالد ے اورووداد تر لک تے می ںک کرای اش علی لم نے فایاجح بت ہش ےکوی 
۱ أم اہن فلا کا ا انی ویڈڑی سےکرد ےا را لوڈ کی شراہکو نہ دیھ کیک کا کے پعدوداپےآ جا کے لل تاس وھ 
جا٘ۓ اد اک روایت مل ی‌الفاظ ہی ںکرتے دو ال لونک ک ےش کےاسں حص کون دیھے جوناف کے سی سے ران کے او ہہک 
ے( الوا ور موچ شریگ: جلرسوم: حدیتہٰ۴٣۳۳)‏ . 
ذب اپن فلام کے۔ ایا کرد ےک صودت مل یگ ا بج کی دوسرے ک خلام کے اتھاچ وکا یا مم 


1 












[ فیورضات رضویه (بڈ) 
دہ ےکیصورت میں ریم اط رق اوی ہوا ”وع لوڈ یکاہ لئ اگل تام سچما جا ہداس حدیث سے مہ بات امت 
ہوئ یک جب ا اون کاو دیا ات راس کےیٛ مکی اس حدکو اترام ہوگا ناف او راو کے درمیالن دتاے- 

ہس ہارے میں حفرت !ا مال ماوعطیفکا کک مہ ہ ےک میا ہدجانے کے بحدلوڈی اپ 1 یقن م ای خر لڈی 
گا ما نمو جا اورک اویڑی ےج سے ستورح کیل ادا کمچ رت ابوسعدک ردای ت کشر گر چکا 
من جضرت ما ش ای فراتے ہی کہ اوہ9 جانے کے بداو یکا من اک مکامستو رہ ) مردکےے تی ماندے 
دو کے ال فقکی بڑیکتابوں میس مرکو ہیں ۔ : 
مصنف نے ا سکی زوس رکیل جیا نکی ہے :آ شارت ہرحالت ‏ طال ہوگی ہے ا کی وہ یہ ہے :ال ےق 
کو فکرنے وا یکوئی ےی پل جال - : ٰ۱ 
7 زادبو یکی عست کے دورا نر ےنا ںگاگ ۱ 
ہین تروع نعل خحرّوَِیٰ عون طقِ لی ز قب لَميَجْزعنةاِیْ 
عینقة رَیممۂ الله ء وَج ِنْکمةا4 كم ھذا لیس بََِوَوٌجعَلَيْهَا وَمُوَالمْعََمْ 
ره ر علت لا يََرَرَخ عَلبع کم نٹ بہت ابی عیقة رج للا آؤٌیگع : 
لْحْموباقِ ون وَجو اکا َقض الاگام لی الع اخیباظاء لاف الین 

٤ك‏ المَفْضُوٰهَ انل یذْجِل عَیْرََا فِیقَسْیقَا ۔ 

تجر 7 ک 

_گرکوی سآ زا ید یکی موجزوگی مس کن کے تر شاو یک لاہ و زاد یگ طا کیا وع سے یا طلاق بای وج ے 

عدت ام رکررقی ہق ا امامالوعلیفہ کےنزدیک درس تں ہوا" سان کن دیک دست موا سا لک بریے'ے " 

ارت پِفاںاً ریس بای باتقرمتکاباعث ہے۔ یا وجرہے :کرٹ جم اٹھان ےکنا لکورت پپ ہیں 

لاقےگاتذددائن کے ذر لیے حعائ ٹیش ہوگا۔ ۱ 

ام لولی فک ول یہ ہے :آ1 زازگورت کے سات یا 'عرت می ایک انقبارے بائی ینک راس ب ےش اخکام بات 
ہیں تو خرانع تام اعقیاط کے پٹ نظ اتی رےگ' یی مکاجم اس کے برخلاف ہے کیک داناصل مقصمد یہ ہے :دوب ری 

عورت ا لآ یم( باری ٹیش دافل یش ہوگی۔ 








ر7 ۱ 














[ قیرضات رضویه (بلڈ) ۱ تشریحات مدليه .] 
اون رک ےک عرتگزارۓے ۶ یس مرا ہب الع 
.ملا رکا کش آ سا ر یی شا کا قول اک رل 02080" کے فراچریشت 
الک نشی الد تھا شنمامیا نک رن می ںکروہ ی٥ک‏ الشعلیۂلم ےپآ تمیں اوران سےسوا لیک یاک را کا ناوند اپ بھاگے 
ہوے خلامو کال کر نے یل اورجب ووان کے قریپ جا چا قہوں نے اک کرد کیادد اپ ماندران منوخددو ٹل 
پگ جا کیک میرم خاوخنے ھا ککیت دال ےرم یں چو ؟ددا نأ یک خی مل لعل کرنے 
جواب مل مایا گی ہا لآ پ جا اتی میں مق یس وانپس ٹیا ورای کرد یا پر ہیی انہوں نے یھ بلایا:یا پچ جھے یم دیاء یل 
وی تہ دوبارہ ٗ می لی العلیہ لی یلم کے سان ھ۱ یی کی اش لی: یہ کر مانے گ کیم اپ ےگھ یس یہن یکیتہارعدت 
۱ خت ہوجاے۔ 
ان اکپنا ےکی نے ان ںگحر پروی دنع ےگ ودج ضا شال عدگ ضاشتکا رت ت7 
ان ہوں نے پجھ سے اس کے علق سوا لکیا اورٹس نے ای بتایا تانہوں نے بھی اى یک پچبرو یکر تے ہو فیصلمکیا سن 
ابوداود ہن ٛسائی ہشن تر ری ہن ان ملجہ: امام تر ری ءائن حبان حا موا دربن ٹیم زج اتال وفیرونے ا حدبیٹ کو قرار 
داے۔ 
حافظائن تک کونا ےک :اس ل1 گی زی وت یک روکرے کب مث ہو سان بی مذا نی اشقال 
عحداوراکا یسا کرام نے قد لکیا۔(زادامعاد(خ 5 مگ 691) 
احناف :الہ مالکیہ کے جمپذزعلاء کے ال ا عالت بی اس کے لیے وہاں سے اتی مض کیا رہ شی ہی ٹل ہنا جائز 
ے؛اوراس کے لیے لا می کرد وت ر ھی ر پاش اخقیا ازکرے یکنردہجیہاں چا ہےز وت ہے لین ش رط ہہ ہ ےکسا دوس رکب 7 
می بھی ووان ا ٛا کی پایند کک ےگ جگ ا ئل کر ادج ثودت اپنے خا نک نگ کے دت انکر رج 
ہوے اہ ما ما تکوچلامتی ہواے دپا ں تہ نی کیکہا کوکش ہے لاد اھ مت الا فکیپارہ 
یکم سک رکیل ابق ے۔ _ 
اس جا پراگ رآ پکا وادروج٘ سکیٹ اپنے خاون دیو گی سے وق ددرۃ گا پال بد تگزارگق ےاددائ کے لے 
مین جن 7 وائیگ مر مںعدےگڑادے۔ 
زا دی جا دلوں ےار مرن کایان 
طوَلِلْحْر/ َْبََرَوَج اَزًْا من الْرائر واقاہ وآ کغ ان روح تین ذِك 
لِنَزڑٰے تعالی وفانکہ: رامَا طَاب لَكُمْمِنْ اليْسَاء می وَنَلات وَ ورک 4ر1 



























[ فیوضات رضویه (بگ)“ 


َِتۂٌَ حَرورِیٌعدۂ چس دہ 

اليْسَاءِ گُکا فی اليّفَارِ .ڑا ) الأیة رقم ۳ من سورة النساء 3 

آ زاین کو یق عاصل ہے :دہ چا 1 زادجورقوں یاکنیٹردوں کے ساتحھشاد یک رسکنا ہے اسے لبیک دقت اس ےزیارہ 
شادیاںکرن کات حامکیڈئیس ہے ا کی دلمل اتا یکا یف مان سے :”ہیں جو ند ذدویا تین باچارخوا ان کے ساتشارق 
راو یتین عدد کے ساس ہونا اس پرزیاد یکو کردا ہے ۔لمام شانیفر اتے ہیں: نأ صرف ای کن کے ات 
شاو یمک رسکی ہے کیوکہان ک ےر یک می اضرددریی ہے اوران کےخلاف دی دوۂ یت ہے جو“ لاد تکر یی بل گور 
منیرھی لو اسم می شال ہوگی ارہ بھی ہے 
تحددازدارع کی مسا لکابیان 

حفرت عا تشد یق شی اوش لی ناف بائی ہیں1 اک لاف اض کے پاس ا لچھی تا او برغ گیا جن سک پرورش مں 
دی اس نے صرف اس مال کے لایس فیا کا ہدام یرہ مق رک رنے کے اس سے ملا عکرلیاشیس پر یت اگ مرا ٠‏ 
خی ہ ےکا برغ اود ال مس بیلڑکی حص دارتی بفاری شریف شض ہ ےک منرت اکن شہاب نے ححفرت علیہ سے ال 

آ یت کا مطلب پر چھا ت2آ پ نے نر بایاہھاےء کرای ترک یکاہ جواپنے دی کے تقغ یی ےس کے مال می ش کیک سے 
اوراے ا کا مال د جال !اتا ہے چا تا جکرال سے نا مر لان جومہردیرداورکے اسے اتا ہے اتا یں دنت 
ا سے عکیاجار ا کرد دا اق غیت وڈ دےاو کی دوس رکیکورت سے جس سے چا انا ا ںکرنے٠_‏ 

برا کے بعدلوگوں نے رسول انڈکی الشعلی زلم سےا کک باہت دریاق تکیااورآ یت (ویستفتونك فی النساء ٤‏ 
ار ال ہوک دہاں فا گیا کہ جب شٹ رلک یک مال دالیا ورک جال دائی ہولی اس دقت تاس کے والی اس سے بے شق 
کرتے ہیں پیرکوئی ون کہ مال د جال پہ ال ہوک راس کے پور ےتقوق ادا نرک کے اس سے انا فا عکک ری :ہاں عدل و 
ناف ے پوداہ :ہق رکر یی کور فی +ورن چون ںکاکوئ اووسی ےص سے ا ہیں اظہارگا ںکرلی دو 
دوس اپے زکاح می ریس اگر چا یں ین جن رش گرا یں ار ارہ یس ےادمہ فا ظا لن دی ممنوں میں ہیں فر بات ہے 
آیت(جاعل الملائکعہ رسلا اولی اجنحتہ مشنی و ثلث ورباع ) یجن فرشخو ںکواڈتوانی انا قاصد ہک رتا ے 
لن ٹس سےبن دودوروں والے ہی ںہ می نشین پروں وا اپنتض چا پروں دا نف تو می ا سے (یادہپر وا لف رخت , 

2 ھی ہی ںکیونگہ ول سے بیقایت شدہ ہےبشن مروکوایک وقت می چارے زیادہ وہ لہ ںکا رن ہے جی کہا لآ یت مں 


: : سال 
.-- 7 تا 








مو ود سے اورجی ےک نر ت این ع اس او جو رکا تقول ہہ یہاں اڈ ھا اپ احان اورانعام میا ن نار سے ہیں رچارے 
ز ید وکی اجازت دی متفورہوقی فرظ ورفربادیاچاتاء : 

حضرت !امش انی رمتد ا عفر اتے ہیں حد بی جو رآ1 نکی وضاح تکرنے ول ہے نے لاد ےک ہوا رسول 
وڈی٥لی‏ اش علی دم ک ےکی کے لئ ار سے زیادہ یو لو ںکا ہیک وقت کرت جا نیس ای پرعل کرام کا جا ہے ال شض 
یںەآل بلنقک /ن میں . . 
.7ں پچییض شی نے کیا ےکرفو ےھ زیا دش کر لی م پچ کو مر نی کو تعدادمقررہے میں +انکااتدلال 
ایت رسو لکر صلی ال علیہ یلم سکیل سے ہے جع اکچ عدیٹ نآ کا ہ ےکآ پکان دی اوءہفادى ٹری فک 
معلی عدیی کےبن راویوں ےگیار ہکا ہے+ضحیت انس سے مردئی ہ ےکآ پ نے چعددہ یو بیں سےہلقرکیا تب روک سی 
بوئ ایک وقت م یگیارہبدیاںآ پ کے پارتیں ۔اتقال کے دقتآ پک فو انیس بشی اڈ کیا اشن , مارے 
علا کرام ا کے جواب مل فرماتے می ںک یآ پکاخسومی تی اٹ یکوایک دنت شی چا ے زیادہ پا رکۓک ابازتنڈل ٠‏ 
ےلیمعضہ لاچ -_ ۱ 

حفرت قیلون بین سل فی تی اث رای خن جب ملمان ہدتتے ہیں قان کے پا ا نکی وی ید یا یں حضو لی القہ ‏ 
علیہ یلم ایشاوفرماتے جن سکران میں ےج یس چا ہوا رکاو با یکویچو دو چنا نہیں نے ایا کیا پک رتحنرت ری خلاطت 
کے زان میس ای ان جب مو ںککجی طلاقی دے دی اوران کو لکواپنامال باضف دیاء ۱ 
ضر تگررنی ادا عزک جب بیمعلوم ہواقھآپ نے فرمایا شایتیرے شیطاان نے بات اچک لی لد رتیرے ول مل 
خال مادیا ا ریپ مرنے دالا ہے ال لے اپنی ویو لکن نے ال کک دی اکردہ تال شہ یی ادراپنا مال اہ ادلادشش 
تقییرکردیایش تج ےم دا ہو ںکراپکی بیدیوں ے رخ کر نےاوراپے اولادسے مال دای لے اکر نے اما کیا تیرے 
تیری ان مطلقہ وی ںوی راوارٹ بنا ںگاکیوگ نے یں ای ڈرے ملق دی سے ادسعلوم وت کت کی نگ بھی 
ا بن ہونے دای ہے اوراگرنے میری بات نہمالی تاد کوٹ پگ دو ںگاکر لوگ تی تپرپھ یی یی ےک ادا لکاقج رہ 
چم گے جات ہیں (سنداح شاف تر نر ان بدا تل یرہ ت0 

م رذ حدیٹ تک انس بپزاوں ‏ ہے ں فرت ری ای عددلا امرف سنداح یش می کن : 
زیادتی صن ےءاگر امام بفاریانے اسے شی فکپاہے او زا کی اتا دک دو اریت تا اکرا ری کی فو کہا یراس 
قیل مر بی :لان ے واللئلم اور پز رگ دن نے بھی اس پرکظا مکیا کین سنداحد دای عدیث کےتمام رادیا نہ یل 
اویشریڈشأفین بر یں ایک اور ذایت یس ہدوت بھی اپ اون کے اتسلران ہو میں طاحظ و( سن فائی) 
۱ ا حدیث سے صاف ا رہوگ اگرار سے زیاد وک ایک وقت می ڈیاح م رکنا جا وت ولیہ کمن سے مینہ 


















8 


شی سا شسا ٹیس انی طاوی د ےکی یں میں تر و 
7 کی و و لے 

حد بی کی حوابد ہیس تج کرد از رمالا پش رما سے پا اںاگرایک سےز ہوں میںعرل واآصاق دہ 

خوف :ون صرف ایک می یر ات اکر اواب یک نتروں سے اتا کرو جیسے ارت ےآ مت(ولن یمر ٦‏ اد تمدل ہین 


کی ۳ وت 


الیےء ولر حرصتم) “ا 
2 لیف ف می کک دوس رت یک کو مضیبت میں تن ڈول 0 ش یادر کو 




























ان5 چس وو اع 
نیس ال کے جح کے تم رت ین اض نے کیا ےپ 







سب سے جوکرے اس نے اج ا کیااور 










2 


ےگا ء جب ول ین اح ہو جا کو 





ول کیو سٌ ا لے ت۔ 
تب رکاپ راد ےک یقرب اہ سےک یت ےچ جا رب م کیا اتاپ( عال ویک ھی 
یت 

نی ایی ترازو ےتا ہے جوایک جو برا ریپ یک نی سکرتاانس کے پا اس ںکانگواوخو دا یا ٹس ے جوا لیس ہے این 
جرموشل ہ کہ جبکوفیوں نے حضرت کن ان شی نعل عن برک قد ابا زیچان کے جداب می خلیق رولس : 
اا ےک ٹم نے ےد اک۔(انی لست بمیزان اعول ) می لمکا تراز ویش ہوں۔ جج این حان وخیر ش٥‏ ایلہف ماد مال 
یق یں مردئی ےک ا کاضعتی ہت لم شک رد 











فیوضات رضویه (طلثم) 





ال وھاقم رح تراغ عیفر مات ہیں ا ل کا مرف ہنا خلا ے ہاں حفرت ا ئک کاقول ہے اسی رع اتولواک بیع ٹل 


یز کرد 

رت بدا بن با :رت حا کش ہنخرت میاہر بکرم رحضرت صن ہححقرت الو ماک نیت الدب ٠‏ 
حفریٹأی رٹ شی رعفرت ٹاک ارت عطابقراسالی نتر تقد ونحفرت سدکی اورجضرت مقاتل بن حیالن دق ہے 
بھی مروٹی ہیں ۔حفر تنک رم دح تار علیہ ےک ھی ابوطا لب کا دی شم رپ کیا٠‏ 

ایام ائن ہج نے ا سے روای تکیا ہے ادرخودامام صا بھی اس یکو پندفرماتے ہیں ۔ بیرف ماجا ہے ای تید یو ںکدان ک ےنپ ر 
خ دلی سے اداکرد اگرو جوگی مقرربد ے ہوں اوج نکوقم نے منظورکیاہوہ ہا اگرعورت خوداپنا سارا تو ابیہتہ ہراب خوگی 
سےم ماگ رد ےو اسے افقیار ہے اور صورت می یگل م روا کا اپ اسقعال یس لان علال یب ہےء مکی اللد 
علیہ لم کے بع دککویا ای لکیاشییبرداجب کے نا کر نہ کوٹ موٹ ہکا نا مىی نا ہو : 

این الی عاتم می حضر تی تی ال ای عنہکاقول مردئی کت مس سے ج بکوئی با رپڑےذ اسے چا کان مد 
سےا کے مال کے تین ددہم اکم وٹیش لے ا نکاشہ خر ید لے اور باز کا آ سان پان اس می م'ائےت حن تن بھلامیاںل 
جائی گ1 یت (ھنیا امریا) ٤2‏ لکورتا داد درس ارک اش کا رحقزت لوا ف ات ہی ںکر لوگ ابی میں 
کا رآپ لیت تنس پر بن یت اق کی اویل اس تنےروک دیاگیا(ائن الی حاغم اوران جرنی) 

ا سک نکرلوگں نے رسولمتول لی ال علیہ یلم سے پو کمانکا برکیا ہنا ا ؟آ پ نے فر ماس جنز ری 
ان کےولی رضا من ہو ایس ( بن الی عا) 

تضو سی الف لی لم نے اپ فل جن م مرف با ود دق ںکا فا کر دیاکرد:اییٹھ ےکھڑے ہوکر چا 
پارسول ال لی اضعلیہ امم ایی اصورت می ا کا مبرکیاہدگا؟ آ پ نے فر مایا جس پہان مال شی ہہ انیس ء اس کے 
ایک راو این اما ضیف ہیں راس می انقطا بھی ہے۔ 


۱ تددازوارج تلق الام ینظریات اورجد بتزیائی افکار 


دا وق سک کشر تک علت بین اکا یا بی ہد کین 
سکیوں دی ہے؟ ال لکی دو ہیں۔ “ 
1 اتکی بن( دو کے ہلت ) ناد لے۔ 
2 مردون کے مقا ےش ا نکینھری یپ گی ہو ہیں۔ 
یقت جکیثودز لک رذ یت مردو کی مر کک ہوئی ہیں ۔اعداددشار کے ماق یرٹ شر نر دس حا ے 


میں ٹیر می بیو وکورٹ موجود ہیں گور تک یئ ال کے لے بہت دشواراورانسرد وکر نے والیچز ہے نی رشوہرداکورتیں میش. 























[ فیرضات رضویه (بلٹ) 
ش یک نی کےا ظا راقی ہیں اورا نکی پیرکی ز نگ اتظار کےکمرے می کر اتی ہے۔ 

آ خرکیابات ہےکہ بڑنی ذمت دجحنت سے پا ہو ےکھانےمودتو ںکوتھاکھانے یں لط فی ںآ تا؟ ا کیا وج یہ ےچ 
اپنے نل ےکا مکرنےکوکبت و یکا حصتی ہیں عالاکہربچوں اورش ج رکے لے کا بی رقبت س ےکرک ہیں ۔کنواری اور یو وکورجیں ‏ 
ریادوھ ای دن نک بے“ متصد اور بددٹی ے' ےزارلٰؤں_دوتول اورت رات دارول کے یہاں شو پردارگورت نکو دک گرا نکانے _ 
اصای مزیبڑہجاجٛے۔ ۱ ا 

مل او راک دگورتو کاعل اسلام نے تعدداز دا کی صصورت بی ڈکالا ‏ ےک سور لکوبیقی ہ ےکا دی شد1مرد کے مات 
اد یک کے اہن رر وائی اود دی رذ یں جات عاص٥‏ لک ریں۔ : 

مردوں می سقولی لکی صلاحت اوریی خواہ تقر ا یشہباقی رق پلننوریں با سال کے بد د پیا لک 
صلاحی تک وٹٹفھتی ہیں ۔ اب جس زان مم کور تک صلاحی تشم ہوجائی ہے مدکی شہوت پا یھی بیدارراقی ہے۔اس لئ اگر 
مردوں کے لے دو رک در یراو و اتا چا کا مخلب کی کے ایک جم روا ا صلاحیت ے 
فاحدداٹھا لکن ہوجاۓےگا۔ 

ال کےعلاد1بہت یئور تم ہو ین میاں تید ےآ عب تک نا سے جدائویں چان اورا رد 
کےاندروجودقرزنداور پا ےم لکی فی وا ؟ شی موجودے ای صور تکس جر می نا ہر د درگ ولا رک خاطرآ نی 
رت میں جلار ہے ادراپنے مق دآکیوں ن حاص٢لکرے؟‏ ۱ 

ایک گر وین بیو ال شو ہرک وی شاد پر" ای کےجنوان سے ماپ رگج متا 

کل لہ کے بعدایک م انی جن توق ںکو ن ےگراان کےشبررش تکی عدالت می حاض رہواادرھام سے خوا پش ک اکرش 
یک لڑکی ےب تکرنا ہوں یراس سے شاد کا جازت دگی جائے او مرا موجودو ید یاں ال بر راشی ہیں اورلل فک بات بے 
ہ ےک ہجو ںگورتقوں نے عدالت کےا مئے ابی رضا من دی کاا ہا رکیا نے حدالت کے ساسئ اپ یجیوریی ا ط رم بیان 
کیک میری تتوں بیدیاں پا بے ہی یکن زراعت کےکاموں من می رات بڑاتی ہیں اس لے ان کوطلاقیبھیآئیس دینا اتا ادرچاتا 
ہو ںک ایگ اوولڑکی سے شاد یکروںاجٹس سے میرے بیہاں اولا د پیا گیا نےجھی ارد رشت کے نام ار ےکہ اک مارا 
ہونے دالاشوہرہمارے دیبات سفیرکپلید کے بہت ایھے لوگوں میں سے ہے ۔ اس کے علادہ ہمارے دیبات جم دوہرار 
عو اورصرف سار سومرد ہیں مردوں می بھی7 رھ یں سےسولہسال کےلڑ کے ہیں شی ہمارےد ییبات یش ایک رد کے 
جھے مس پا عو رق پڑنی میں .ان د لال کے پٹ یف امیس چچٹھی وید منوںق جا ےجب کی ہے۔ 

جوقافون سردکوا سک خواہش پر نکرنے رےنیشنی او دکی خواپ کو پودی ند ہونے دے 1کیا دومرد ےت میں نام 
تانونیںرے۔؟ 


ے ٠ے‏ رت 









[ فیوضات رضویه (بلكٌن) 


علاد وکون سااییا ام ایق ےکموا ارے مس کل داع نرہواوڈل کےاندراون وتڈازن موجودرے؟ 


بیایگ دوگ حا لوان گی اضردرت ہے اور ایک وی یقت ہے ج سکاسا مکنا ھی ہےہ یگ اضانہ نی رے۔ ' 
ابیطرح اگ ہوگا کنا ےک ود ت از نان م از خ کیاکی رگرتار ہو جا جوۃ ا علاہوادیستری سے ۱ 


اک سی شوہ دوس کی طرف عردیٹہوتے لکو کی نہ ہواوراسلا عقت و لاخ کیخال فکا مکی اجازت دنا ایل اپ 
دوس رک ا شادیکیگی نوک در ےق یکتابداش م برگا ۔ال۸رق پقدرازراع کے نون سے مہجرکون سا طربیقہ ہے جس سے مرگ 
ضرورت وی +دجاۓے؟ 

ایاعر اگرش بی اڑی یناریش ملا ہو جاۓ جون قائل علاحع ہواوریسی راہیشعورت کے لے نقصائن دہ ہوتو الکو" ۳ 
ہ ےک ہاشمی ا سلا مکی مرف نج کہ کے طلا قکیخوائل لک ےاورحاک شرع شوہ رے ا کوطلاقی دلوا ےگا ۔اگرش ہرطلاتی 
دیےپ تار ول ماش ران اقترا تکواستعا لک سےخو رطق انز لگكاے_ 

بالگ سودت مک جب ثودت زشم ہنی ما وکیا یہت کردا یلا دید ےاررا کضزجل ے 
ڈرلیمعام۔ شرے کے بیس روسا ما لووں میں ایک اودفردکا اضاطکردے؟ پاچ رتعدداز وا پک کرت ہوے دوسرکی شادگ یکر . 
ے اور ال گور کاپ کر ہنا ٹس رکرک حا وسما پیک ائے؟ ا نے دو ۶ یسور ت ہت ے ینک نم٠‏ سکورتہ نے ان نگ 
کےےتی تےکوٹوہ رکےگھ ری گزارا وس کے در خوٹی سرت جس برابرکیش رک دی ہوکیانصراف اور وجدا کا تقاضانے ے 


اس سم سو مت ہا ہت ۱ 


ے٤‏ 
اعت موی دی بے راودو یکا درک ا مگرنے عی کے لے اسم نے تعددازوارع جیما موڑ قانرن ایچادکیا 

ے* نس سے لاکھوںمورقو کو اکرافات' تنس سے ناکرا نک فطرکیشورداولا کی خوا؟ کوپہراکیاجاسکتاے۔ 
ری یی یں جبکردڈوں ارول ائل من مار یہ کی وش افش برکے ری مو ںی ان نے 
نٹ کحکومت ے بین کےاندر تیدداز واج کے قانون کے فا کی بات ککی ان یسا کی ناش تک وع سے ا نکیا انگ پر 


نمی سک یکئی اور خو یا نے ا مت کو یم تیم نویس فی کیااس لے کو رت تقاف اخلاتی مفاسراورأٹی بےراورو گا 


گار ہوککین ا ودنا ولا دک یکا رون 
نندداز واج مش ری اخبارات ےگڑنے 

در عالشکبر جک کے بعد جیش کی بے شوہ رعورقوں نے علومت سے تعدداز واج کے انون کے نفا کا مطالہکیا کہ 
ود ںکی شر وفطری ماک( ش پرداولادِ اس ھت جن سکا تی ہداکہ پودایورپ بدکادیکااڈامن 


ام یطرزاگودقو کی صورت می جب رد دوثورت دونوں کے مصا رح رر کے چا میں تعدداز وا عحکیاصورت کے ۔ 


إ۱ 

























فیوضات رضویه (طلم) 
گیا زندگ کی وش تما ہہ د.د سد سنردوں ‌اوگرروں -' 
کی زاد بھی ئورقوں کے ول سے( شوہ ر) کی خوایشٹ ینس دو لی .کم بھی بعت جوا ین ظریی ای نآ دم گا تلاٹی ہیں۔ 
خاما مکی صودقوں اورترقیوں کے پاوجودجواتھا جڑشی کےاند ول کے لے ہیا ا گی گودرت اپ طاظت ر 
پاصدارگی کے لے ش9 پرکی 72 سی ہیں ٤ے۔‏ 
مخر بکاوگی ےکہال نے گورقوں کے سا بڑکیاعہر ائی ری ہے اوران کائلآزادیچٹی سے۔اگرایا انی 
چائزخواہٹوں اورک سان کنا کےسا سم ےکیوں د موا رکٹ یکرت ے؟ ا نکوان کے اسک یف میضے تفر خد وت وت اولا در ے 
کیو کر مکرتاے؟ 
ایک مرد کےگھ یس ایک باچنورقوں کے س اتھکر نکی کر نے پآ مادگی خودجاتی ےکہ پش ہرک ادرتائی گنن 
سے تعدداز اع بہت ہے۔ یہ بے چپاددمرد ہے جو شادیا کر کےا ذمددار یوں مل اضاف /لتاے- ‌ 
ایک پھواکھی معز غاقن جنہوں نےطزق ڈاکٹی کی ڈوگری حا لکی ہے اس مل براظھار دا ےکرتے بدئۓے 
و الفاظط رٹ رسکی ؟ ہیں :کو بی عورت چا ہے دہ کہ یکاہ یا دوس رک کول اور تعدرازواع ےا لکول نتصما نل 
ہوتا الہش وبات بی ہ ےک اس قانون سے مردو ںکوضررپنچھا ےکیوکلہا نکا اوہ ہڈہ جا ا ہے ا نکیانکلیف زیادہہ جال ے 
ال ل کہ ج بکوکی مردسی عورت سے شادٹ یکربےگا وش رما ء خلا ق اف اورم :کور ت کاڈ مہدا ہوگااو رآ رع تک ال 
عورت کے شابان شان دسال زنرگی مہ اکرنامر دکافرمیضہہدگا۔ ای ط رع عورت ک یحم تک ذ مددارٹ چیا پہ وگ شش بیارل 
کی صورت می علاج معاپگرانااورال کے مصرارف برداش تکرہوں گے اورخطرات سے بچانچھی ا کا خیش ہوگا۔ 
مدان چڑیں می کوتا کرجا ا عرف ا سکوف ران لک انام دی پرجبو رک ےگااس اون کےقیرے کے لواطا سے 
تدداز واج ےل یں نا واضۃ جیت اتا چودقو کی زان سے ہوتے میں مرد ریت مردوں کے اتا ہیں ج وت ںکی ۱ 
زان ے ہو بے ہیں .یو رٹیں وٹ یکی ط رع در کم ہ رجہ ال را گکوالا ہق رلقی ہیں( گو یاہیگودت لک بے وق نی اورمردو ںکی 
عتل مندی ہے ) کید درتقیقت مر طف تمہت بی اکر کے شاو سے دو کت ج ںیو ا قاخون سے ای سان ے 
عورقو ںکوکئ فقصانکئیس ہے اورمرد یہ چا ہت ےکہقانوی پاندیی سپ کراپنیگسی خوائش پور کمتار ےگ نادان قورت ال < 
با ت کی سکجھ پانی۔اگر اریم رد ددیدیاں یں بھی لن ےکور تکوکول نتصا ٹس پٹ روعائی طود پزگور تکو یا ضا 
بھوتا ‏ ےک یر ےش ہرکی ددسری ید یھی کن بر دحا تحلی بھی شی کیل ہے۔ کرد کی کھائی ہوک با نے اور 
ان لک دی ہہ ےن ماشہء سان می لوکو ںکیکئی بویا ہو ی تی ا ببھی ایی الیل جای کرای کگھ ریم دوجو یویاںل 
ک نگ کر ہیں ا یکوس ا کوک لیف ٹیس ہین مردوں کے بیکاے می کراب ا وی یف کا سال 
ہونے لگ ہےاگرواقعا دوسریی چیک باعحٹنکلیف ہوٹی فو پیل زمانے ٹس میاصا کیو ھا؟ 





فیرضات رضویه (جل) 








بآ پٹکیفرب نے ش ما ددار دا ائرقر رر ےد دی خوہل( شپرواولاہ) جس 
سام وکو لاعت لآ رادید چا ےا وی7 آادگی جومصارغ فردیااشتاع کے لے نقدان دہ وہہ کسی تت ‏ : ایازیڈں ٭ 
ریا ٠‏ 

چوک اسلا انرم عدل وانصاف فردواا کی سعادتکااہم جزو ای لئے تحددازواع میس بی اسلام نے 
عداا تکیش گی ہاو ریف امور شی ئودرقوں کے ساتم کی عدالت برقی جائۓ اس سلیل میس ققہ اسلائی کے اندر بہت زیادہ 
دستورتائۓ گن ہیں اد وت کی ابر کےنقواق وخ ہی یہ ند وط رق ےنات دی ے۔ 

بتک انی عو ری گا یں جودضاورفیت کےسا تاپ ش ہرد ںکودوسرکیشاد کا جات دےد بت ہیں یرت ںی نے 
رض منداال جا تکی ول نخ کہ تردازواخ کامظل اما ارت ے مآ ہگ ے۔ا گر یخلاف شر قاخون ×7 
عور تی بھی قبت پرمروگور دوس رکا شاد کی اجازت نہب گان 

اکر یگھ ری ج رخضگی٠‏ ؛اختافات دکھائی د نے ہی نذا کا ضرف ہہ ہ ےکہردہاں اتیاز بت جانا ہےکورقوں کے ساد 
انساف کی :دنا ہے اسلاممکااعلان ہیاوراگرشیوں کے پارے مس انیساف نکر س کا خطرہ نہذ جوگو تی ہیں بین ہیں دوجین 
نادان سے کا حکراواوراکراان شی بھی انصاف ن یکاخ مرف ایک یاج کر ہارنے ادگ کیت توبات 
اا٘صاف ے: تیاوزتکرنے حتەری ب7 ے۔ 

فقمر یٹ اوتوا کے رو سار و سم سو تا 

فریفریش بیویوں ے انتصاف کر ن ےک وج ےگھ یلد ماحول مہ روحبت کے جیاۓ دکتاہواش نم بن اتا ہے۔اس لے سلرانوں 
کے اخا لک طرف تاجرد پیر اعلام کے اکا مک گرا یکو چنا اب اک یتقیقت کا پت گل کے ۔اسلام کے ا ندرا بھی 
گر دستوروتقانون مو جود ہیں ج نکی ہناءپرمردو ںکوگورتوں سے منصفانسلوککر نے پرزورکیا جا سنا ہےمشل اگ رکوکی رد یئ یکا نان د 
فنٹڈں دیایامو ںی عدالت ےکا وی لیتاداپی اکا صائ پش کرت وا ے شر با ہگا وم کومز 
ل نیدی جائےگی۔ 

نہد پا ڈاگی جھکاوانا نک قزرت سے باہرک جز ےاوربہیانن ہ ےکس یورت کے اندرزید حوفیات ہیں 
جم کی بناءبرعرداس سے زیادوحب تکرت ہو امی لے اسلام نے مردکوان وفقہ مکان ٢‏ پجستری اورتمام روعالی ؛جسمالی اور الی 
خوابشا تک مساوات پرد ڑکیا ےلژنی جو زی انسان ک ےھ کی ہیں ان یں عدالت ش رط ہے اس مم کمن مکی زیا دی اوزگرو 
تم چائونئیں لکن جو بات انسان کےا سے با ہیں انم عدالت شی ے۔ 

عودوں کے لے جن تقو نکی اگ زنری یس زیادواہیت نے اسلام نے ا نکی تطاخش تکی ہے ادری شبات ےکم 
دلا ا وک و سےاگر رتا و فرق جا ےب حور ت کے توق ضائع ہوتے یکن اک ری قورت ےنیل ہونے کے 















ادجود با راک ہکان :اور رود ت زنرگی میں ۱> تر وفی یکول فرقائیں پڑتا۔ ما عدالت کہ دا کام 
رت از برا ری نان یکو ابمیت یں ہے ۔ائی لن نا گی ز نگل یس بےہ راکآ جاڈییس چا ×دنے دنیا مان ۔ترآن 
کا یثورت مق( یش جردارد پش ہر) کرادت دز ندگی کے ےی مت چنا اتی کی مو نہیں 
انا ہک ید لوں کے اھ فی ت پیٹ ںآ نے اود نکد نچ باریس کچوڑ دے۔ ٰ 

تورم رکائما سک مانے مس جب اکم :ذذ ات جن اتخاب کے پای چاد دبا ںای اناگ پان تا گار 
سب کے اتد انصماف شک سذ صر ف ایک یدئی اکن ذاکرداوراک رانا بھ اکر کت *و اد ید ہو سے یاد ہیس رھ تا : 
ارم کے ذری اسلام نے تندداز داع کے نی رمادلان متا ڈودلاں کےححق سے لا پہواجٰ اوزشقی انان تی کا 
دیپ پا دی مائمرکردی اود ہزم تم کا یک ردیا۔ 

ملمالوں یں جو ری نفانون کے پابند تھے ان جس الیک لو کبھی سے ہیں جنیوں نے مورقں کے مرنے کے بی 
عدالت وانصاف کے دا نکو اھ ےی س تچ وڑ اش 

“از بن تل سحالی برک ددجیدیاں“ نی اود ظا اون یس دولوں ایک ہا تحدفزت ہہونیں _ موا زی اطلرعنہ ربقتگی 
عدل انصاف ےکام لیا جا جے ےکی کو پل نکیا جائے ۔ چنا غانہوں نے کا کے لن جانا نیا سےکا لیا 
تعرراز وا نج ٹٹل' اضر ا ہری ناکرا کایان ۱ 

مغرب می ںکھیٹن,ض ای منصف واج داش مند چدا ود ئے ہیں جنیوں نے کان غورد نوتس کے بعد فیس دیات 
مہ تحددازداق معاشر ےکی ایگ اہ ضردرت ے۔ 

مشپور جننوفسفی شو اد( 0 90۳1006111) اٹ کاب گورترں کے بادے بی چن اف مکی یکرتا ہے : 
جس رہب میں تعدداز داع کا قالون من جود ہے اس یں ا کاامکان ہ ےک نود کی ایا کٹر: عت یگل کےتریب +شہر 
ہرذ داوس پیست ے جنکنادہد ین لورپ کے اندرلیسا ماس با تک جاز تل دییاال لے شو پردارگور پیش چر 
وا مررتژں ےگ یگزاکم داجس ہیں۔ بب تک یکنوار یں شو ہرک یآ رزد ل ےگ راود بہت کی وٹ اولادکی خواپٹل ت ےرا دیا 
سے پل یں اور جب ت سی ٹور اورل کیا نمی خوا کش کے پتھوں بجبود:ہ کرای عذ تکھوڈٹیشعیل او بدنامہ وی اورساری زنر 
ہیں وتھائی می چلتی ر ہیں اوراغا مکاراپی فطرکی نوا ہش تک نز کی اگرتعدداز واج کا قانوان ہوتاقري بات دہولی۔ 

ال خور خوش کے بی یکوئی دیلی یک سی مر دک تدی زم نکیل کرو یا نمو ا لکل دع ے 
عا وق دہ بے اد ود و یاثورت سے شاد یکیوں شہکرے؟ ا کاجوابلی اود یا چا ریسا کے پا کک جوا نی ہے 
زین ادن دو ہوتا ہے جس کےسہارے( ند یکی سعاد تفوظار ہے ضہکرد وش پک بدوات زی مک موندین جائۓے-۔ 
آلیسٹ 80۳00 ۱۸۱۴ ) تر کر ہے ۔مخر بکالٹوئی ‏ ےکراس نے تحددازواع کے تال نی تو لکیا 











[ نیوضات رضریه (بلك) 


ین داقیت یی حک راقو کے بیقافون مخرب مس موجدہنے باییمحیکیمردجب ای مو تہ سےسی رو جا تا پت کہا 
نان اد دی بی ادا وچوں مل مارک مار پر ےکک پہا اشن ا یکئی ذح دای چسویں یی کرتاو کور ت کے 
حالت رارد اکور تک حالت سے بت ہے جوا نون شوہ ری سے بال ہے والی ہے نادان شوہ رکے مامت زندگ 
کرد ہے۔ یی جب برارو ںگوق کورات کے وقت رڑگوں پرج ران گر داں کھتی ہو ں7 جو راسو نی ہو ںکرا خرب 


کواسلام کےتحدداز راخ کے نوا پ پرگزا تر کی سکرنا چا ہے ۔ جوکورت تددداز واج قانون کے مات ش ہررھتی ہےہگود : 


می چو تھے یچ ری ہے او رایت اترام کے ساتھوٹوہ رکے انان یں زندگ ہس رکرتی ہو برا ول زارد ال 
عورت سے بہت ہے جوگ کو ج ان وپ ینا ںگھڑتی سےہگور میں نا چا ئز بر تی ےجس ہ ےکی ا نوٹی ایت خا ال 
یں ہے جودوصرو ںکیشوقوں کےقر ا کاو پریعینٹ چ بجی ہے۔ ۱ 

ڈاک کوسشاولیون (801 2ج 81097۷ .0۴ پگھتا سے ۔شرقی دم درداج یش سے تعددازواع کے تن ےک 
مغرب میں جس فد رف اط ری سے ٹن لک یاگیا سے“ ابی رم کے باارے می ایا ایس ہواہےء اوس بھی“ سے بمخرب نے تنا 
لی کی ےیٹتئی تعددازواج کے مت پک سے ە یی داقعامفیرہوں اور یھی معلو مکرہشرقی می تعددازواغ کالہ 
مخرب کے فرجیاازدواع ےکم مر کم اراس م کیاکی ہے ۔میراق قد ہےکہ تقعدداز داع کاشرگ مل برلاظ 
ے؟ہردشاکستہ ہے ۔(امانی اضیار رد تفص نی رکز اری فان راططاعات :ُالبان تن اسلام رب ) ٰ 
فلا نس نیک وقت ددےزیادہشاذیا ںی ںکرکتا 

برَمَجْرز لِنعَد ان مَرَرَِ این فّ4 زقال َيك تَمُزز1فییٔ عز 

الیْگاج بِمْْنَة الکو ِنكۂ تی ملگۂ بر اذ العولی .ا ا الرِق مض فَترَوَعْ 
تر جم 
ظا کے لے یہ بات جائنڈکیں ہے :دہ دو سے زیادو خوا جن کے ساتحھ شاو یکرے۔امام ما لک علیہ ال ریف مات ہیں :ال 
کے چارشادیاں کناچا ار دای کا ہہ ہے۔ کا کے اخقبار سے وو فلا م لن کے نزدیک؟ زادمردگی ما ضر ہے جا لک 
کردہاپتے 1 تا کی اجازت کے ہیی شادیکرنے کات رکتاہے۔ ہماری ول بی ہے ۔خلائی (ٹھتوںکو)ضص فکرد بل ہت 
خلا ددشادیا ںکرکماہے اور راٹس چارشادیا ںکرسکتا تام دی کے شر کو ہکیاجاکے۔ 
آ یت تحدداز داع سے امام شا کام ریف ا تدلالکرا 

حفرت اما شی وا ای ہن تی یش ادف تل عنسےداوی تکر ت ہی ںکرانھوں نےےفر مایا" :غلام دوورقرلے 











/ 














فیوضات رضریه (جلام) : 
یا حکرسکتاے؛ز یاو نیس ۔( مل ککہرکی ؛کتاب النکاغ ہل الند مٹ۰ء۳۸۹2) 
مضرت ام ش انی یہ الرم نے منل یڑ خلا مکی دوشاد یں کے جوازکا اتد فال ا ںآ یکر بیس ےکیاہ کرس مج 
چارشاد یو ںک اباح تکاغ وت ےا نک ول اوراتندلای ہہ ہ کہ چارشاد یو ںکیلےمردی مال طوداوران کے دی رکفالتق 
ملا می خوکل ہو کی صلاعیت ہوٹی چا پی امم برصلاحہں یں ہوقہس لے ا یکپ دشادو کا جات 
ہے۔ا را حا فکا اتی رت بی ہاور ہم تحضر ت امام شا نی علیہالرحم ا کی دیمل سے انا نکھت ہوئے امن نان 
ا .کیل ےیں۔ -- 
قال الشافعیٰ :قال الله تبارك وتعالی :( فانکحواما طاب لکم من الیساء مٹنی 
وشلاٹ ورباع فان غتم الا تعدلوا فواحدة او ما ملکت ایمانکم ) فکان بینا فی 
الآیة ( واللہ اعلمٰ): ان الممخاطبین بھا :الأحرار لقولەعز وجل( فواحدة اوما 
ملکت أیمانکم ) ( لأنه) لا یملك إلا الأحرار ۔وقولہ تعالی :( ذلك ادنی الا 
تعولوا ) ء فانما یعول من له المال ولا مال للعبد ۔(احکام القران ؛ ص۱۸۰ ءشافعی) 
ء‫ ححضرت امام شا نی علیہ الرمہ نے مرکو ہآیت مبارکہ سے یرامقدلا لیا ہ ےکم دو دواورخ٘ن :ان او ریا رکاگە مآزار 
وو کی کیک لیذ کت ھت رام کے الک یں رتا سای لے ا انم نکی 
شہوگا۔ . 
نی جو یکوطلاقی د نے کے ابی شاو یکر ن ےکابیان 
قَال وو ےچ در ا 
تَعَيیَ یك وَفْه یِلاث الشَافْعيَ رَحمَۂ 


احْت ۰ 


١ 





ہم 
فرایا:ا 7270 زاس ار یں سن ا نان وی اد نی شاری 


1 مہ سی وت ا لکیاظیر وو مل 
7 .و سرت سو وت 


7ے تھی ات 















فیوضات رضویه (لمم) (ددے 


بای نا ےک مات٤ایان‏ 


علامما: بن 3را 





ری علیہ الرح بح بج ا نے اق چ می نید یکو الا رتقی دئی سے 
طللاقی ہاو خلا وکرا مک اک ہما ےکرعدت کشم ہونے میں ر+ تی طلاقی دالیکورت یدک یت ر ہی _ 
۱ وجب بپثايت ہوک یکرائج نک دہ پک تدئی ہیا پ کیم مس جو جا ہےک یع رکرا ء۷ 7 
زایٹ کے لیے ی اون کہا ے زیر یں رھ گے تق ایک ہی وقت می ووسب ا 
یل مند دج ذ بل عد یت میں یلق ہے :ای نگم شی الہ تھا ی نایا نکھرے جیںکفیان نل شی رض بھی عد 
ملمان ہو جا لیت مل ال نکی و ہویاںٗ یس جوان کے اج لان ہوکفیں تو یرم مکی اہ علیہ لم سےا تچ ویک 
( ااناشش سے چارکواختیاکرنے ) س7ت زی مرمۓر( 1۹29) : 

مندرجہ الا سور سے مدان ہوا مرد کے د کے لیے ہی چان زی سک ودطلاقی رج کی عافت می پاچ یی سے اد یکر ےہا 
لی ےکہاک رر اک نے پان خورق لکوت عکردیا۔ 

می پرکرام اور ما رع اورسمارے ایل ستت علا را مک قوی اور“ ری ھا ےر بھی مرد کے لیے اپنے ناش 
اتد یں سے یاددرکنا انیس جرف نیک ریم سی ال علیہ یلم اس سے فی ہیں( مفتی لن تام( 7/104 ) 
زناکے ٹج بیس عالمہہودنے وا یگورت سے شا د یکا م 


َال وین تَوَوَج یلین رن جاز الیگاخ رََبَكزقا عَنّى تَسَمَ عنلمَاءء وَهذَاعِْة 


و ا ۰ 


مُحَمّد .وَقَال ابو یُوْسُف رَحِمَۂ اللہ :لاح قایڈ <وَاِن گان الْعَنلُ 


















آىیٔ حَی 
َابت التَحَِ فَاليْكاح بَاطل يالإجْمَاع >3 ٢‏ 
ئل يِمرقة لْعتر زا عنز َ1 
رََقْمَ اھ ین الْمْعَتاتِ ال وَُرتة وی کیل يَسقیَ ما زز زع قرو 
وَإلاميتَغٌ فی قایتِ اَم لِحَق صَاجپ المَاء وَلَحْرمَة ِلڑانی ۰ 





بُوشف رَحمۂ الله او امْنَاغ فی 






.5 


تهُلا جِناَة ین ء وَلِھذَا لَم يَجْز اِنْفَطة 


رہ 

فر ما ارک ینف نام سے تج میں عا لم ہونے وا عورت کے ساتھہ شاو یکر لے و وہ لاح درست ہوگ' ا جم سردال 
عورت کے س اتال دق تکک یی کر ےگا جب کک دوجورت بی کشم ضددے۔ یگ کی امام اوضیقہاورامام شھہ کے نز یک 
ہے۔امام ابو لیسف فرماتے ہیں: نا فاسدشار ہوگا۔اگر وہل ایت خلصب طف کا بالا ما باشل شا ہوگا۔ امام 














فیوضات رضویه (بلاٹم) 
ابو لیس کی ولنل مہ ہے :ال می یت کن ےکی نعل کی حمت ہے اود یتم ر: فائل اترام بے نکاس ےکوی جم 
سرز نٹ ہوا۔ کی وعہ ہے :ا سےسا اکر نا جائزیس ہے۔ بجی ای نکیا دی مہ ہے :ای غدرت ال گودقال شی شائللی ہے جذمس 
کے ذر یت علائل طابت ہہوگی ہیں ۔ وی یکوترام اس لےقرارد گیا تاکردہ اپتے ال کے ذ د یٹ ددسرنے کےکھو تتکوسی راب نہ 
کے اب م خاش شش ےئل کم صض ہیاس مت کا زناہکرنے 
وانے کےسا ایامک ہیں ے۔ : : 
2 7 
الزايیٰ لا تک لا زم اَزمُنْرِكَاً َ لیا نت لا زان آڑ مغ و 
خْرْمَ ذِِكَ علی الْمُزييْنَ ۔زالور:٣)‏ 
اکا ردان نکر ےکر بدکازگورت یا شک دالی سے اور بدکاگورت سے نکاح نکر ےکر بدکا میا اترک اوریلام 
یمان دالوں پرھرام ہے( کنزالایمان) 
صدررالا نال مولا نام الد بن مر دی علیالر کھت ہیں ۔ برا اسلام ٹل زائہ سے شیا کنا مرا تع دش 
آیت 'واڈیککھواال ام نم 'سےمنسوغ وکیا۔(خ زان الھرفان بوں۳) ۱ 
زا اوران کےا کے بارے رت ا+ام 
عافطدار نکش کھت میں ےا و 
ال بر ےکا لویب کیل ج بیکارت ےپ وت چا ھا نشرک ہووت )اتال 
نیہ ہو۔ 
این ماس ری ا تتاکی عدرے یسنج مدکی ہ کہ یہال ٹا بے ما ادمائے“ نز اغگارت ےڑ: کاریا ارک 
مرددی ز کرت ہے .یی اقول یا گرم سید جیرعروہ دن زنر٠‏ ضا کول ہا منیان‌ادریہت ے بنرگ 
مفسرین سے خزدی سے مومنوں پر بیترام شی نا کا ری کنا او اح گورقول سے نار اکنا یا عفیفادد اک دا نگورا نک 
ایےزانوں کناٹ دیا۔ 
. بن عاس ری ال تقاگی عن سے مردی ہ کہ بدکاگودرقوں سے ا کر مصسلمافوں پرتام ہے تچے او رآ 7 
(مسحصتت غیر مسافحات ولا متخذات اخدان) مر وت سن 
اوصاف ہونے چا وو پاک دان ہوں ٠‏ دو برکا رن ہول> نہ چودکی چیچ برےلوکوں سے نے نے 
وف مردوں یں گی ہو ےکامیا نک یاکیاہے- 





نو۲ مت 








فیرضات رضویه (مٹم) 
ای گا 8 ا رمتاشعل یکا مان ے تی اور پاک داسکن‌لرا نکا نا بدکارثدرت ےج یس ہوا جب ت ککدہ 
ق نکر لے ہا بعداز قد نیا درست ہے۔ ای رم بھوک بھایء اک دان :غیغیگورق لکا کا الا برکارلوگوں ے 
منقریئں ہتا۔ جبگگ وہ چےرل سےاپنے اس اپاکتل ےتذ نکر ل ےکیونکرف مان ال ےکی مومتوں پت امکردیا 
گیاے۔ : 
ای یھ نے ا مھ زدل نی ایک برا کرت ےہا عکر لی ےکی ا از ت1 لی اشعلی لم حطل بک آپ 
صلی ال علیہ مل نے مھی؟ یتپ ھکرسنائی .ایک اورردایت مس ےکر ا کی طلب !ات پر ینآ یت ا گا- 

ت خی شریف یس ہےک ایک مال یج نکا نام مرش بن الوم تھا کہ سے ملمان قی ریو ںکوانھالا یکر تے تھے اود مد ہے 
اد ہاکرتے تے۔ نات نال ایک برکارگورت کے رپا کرت تی۔ جالیت کےزمانے می ان کا اس عورت ےتکن تھا۔ 
حخرت م مد شی اللدتوالی عندفرباتے ہیں ایک مرج بی ایک قد یکول ن ےکی ےک ری گیا۔ جس ایک بای دیوا کے یچ 
پچپاراتکادتتتاچا دن چگی ہوگتی۔افاق ات1 کی ودج لی بک پیا نبھی لیا اور داز در ےکرکہاکیام مد ہے؟' 
رن ےکھاال مرشد ہوں ۔ا نے بک خٹی نکی اوھ ےکی چلورات میرے ہا گزرنا- 

ن کہا عناق الڈرتھانی نے زا کارک ما کرد ہے۔ جب دہ میں ہوئی ذس نے بج پلڑدان ےکی ےل پچانا رو 
کیاکہراے شیے دالد ہوشیار ہو جاؤ یھو چو گیاہےں بجی ہے جوقہار ے قرو ںکو اکر لے ا اکرتاہے۔ لوک جاک اش اور 
مہ دی جھے پپڑنے مکل مر رے تچ دوڑے۔ یل یا بن رک ر کے خندقی کے رات بھا گا اورایک طارش جاپچپاد یلا لگا 
میرے تی پچ زار بآ ینم ایس نرلا۔ بد ہیں شا بکرےکوٹیشے ولا نکا پاب ئیرے ‏ رپرآر فان اللہ ٠‏ 
نے ایس انداکردیا۔ ا نکی ڈیا ہیں جھپرنہ نے میں ۔ادع راج ڈحوت با لکروائیل ےئ ٹس نے نھد رکز ارکر جب بی لقن 
کرکیاکیردہ پگ رسو گے ہوں گل یہان ے پا برک ےکی دراو لی اودوہی کٹ کرس مسلمان قد یکواپ یکم رپ چڑ ھا یا اوردال نے 

نے بھاگ۔ چنکدہ بھی بدن کے تھے۔ مس جب ازخرمش پچپاق تن کگیایل نے شک رسے اعا ران کے بن نکھولی د بے 
اور زاوکردیا۔ اب اٹھاحا چلا نا ہے گیا۔ پانکہعنا کاحبت میرے ول مھ چھی. میس نے رسول انیل ال علی یلم سے 
اجاتچایٴ کش اس سے کا کرگوں۔آ پ ”لی ال نکی ریلم خاش ہورہے۔ می نے دوبار می سوا یل کیا ئگ ڑگ 1پ بس 
ال علی ریلم خاموش زہےادر یآ بت !تر یق تضو لی اوٹرعلی یلم نے فر ایا اے مم ذاش سے کا زا امش رک ہیکرتا پت 
السا ےت مکاح کاارادوکھوڑرۓے۔ 

ا ماود داورضیائ یھی اے انی مض نک کاب نام لاتے ہیں ۔ اود وددشیردیش ہج زائی جم روڈ ےنگ ہچ 
جو دواپے یی سے بی مار رکا ے.سنداام امرش ہے رسول ا صلی علیہ یف ماتے ہیں :ٹنم کے لوگ ہیں جھ 

۱ جزت میں نہ اہی گنوج نکی طرف اتکی نظ روعت سے ذ دی ھگ-(۸) میں با پکانافربان۔(٢)‏ دوورش جمردوں 














تی مشا ھی تکگھ یں۔(۳) اورد یوث ۔او ری ہم ےلوگ جیں جن نکی طرف اق توایی نت سد بُھگا-(۷) اں ا پک 
ذفر ان (۴) ب شک نٹ ےکا حا دی (۳) اورازنہکی راومش د ےکر نر اصان جہنائے دالا .نمس ےآ پفراتق یں ٹھنائم کے 
ھی نے جنت تر مکردئی ہے(١)‏ بیشکا شرائل۔(۴) ہو یا پکا:فرمان۔(۳) اوراپ ےھ ردالوں مل 


کی او ھن کی 
تس مو 


وگ ہیں جن پراشرا 








ا 
ا 
أ 





درسئرو! ا انی م کی ا 
اما ام تھی کٹ 


ت کہ یسا 


ت۶ چ۶ ہے سے ھک نی کی ای س۱۸ 








مس بسن سکع لت وم وی ں ماد | 











زگ 3 
سض نے اک ید ماک ےا ذخا بت اخ پ کل یں میا نکی انم تک دب لکا 

اترامہوتاے- 

۱ اکیاکے جواب لعف نے یہاں س جامت ما نکی ے: :ٹا بت لکل می ماع نکی دب لکاا ر۱ میس ہے پا انی 
سک امام تکی وجہ ےاج ا کاوو طف ے یذ۶ رن وھ کے لے اس وعیتکاکوتی انز امیس ہوا ہے۔ 
نا زاغیاکے بعداباحت جما کی بیان 

ال یمارگ ینا حا فا گر چا یدرس ے موا یں 
جب کک دہ کشم ند ے کہا کا پائی خی یکن قکومیراب :ک ے ہیاکیال کہ بماراے عالکہ کے کو بال ات ہیں ماور 
اس ےجود ای نے ہیا کیا تھ الکو جما بھی جائ ہے۔(درقا تاب النکا نل کی عبات )ٴ 

جحضرت عا رہق می ںکہختاین ال دقام نے اپنے بھائی سعداین الی دقائ کو وصین تک کہ ز مکی لوظب یکا ڑکا میرے 
سے تم الکو لے لیا نام کے سال معد نے ا لٹ کےکو ٹےلیاادرک ہلک می را جا ہے جیہائن ز معرن ےک کے 
میرابھائی ہے پمردہدوفوں انا متا لہ رسو لک یسل ی لعل لم کے پا لے نے اورسعد نٹ ےکہاکہ یڈ ڑکا میا بھائی ہے اورمرے 
جا پکیالوفقدکی کا ٹا ہے وییرے باپ کے استز بر پیدا ہوا ہے ۔ رسو لک سی علیہ نے وو ں یا با تک نکرفر ا اکیپد 
انز معراس پچ کےقم جی تقرا رہ ہکیونکہ پ صا حب فراش کی ططرف موب ہوا ہےاورزائی کے لت ےنب درا مدکی سے 

ایال گار گکاصوجب ے) رآ تحف نل وذ لی کم نے حخرتسودو بت زسعہ ایق الاک سے پردہ 
ک یکر دکیڑنگہ اس شی کی شباہت نظ رآ فی ہے چنا فی حضرت سو دہ ان کے کے سات جج یی لآ میں یہا ںک کک د+ وص لبع 
ہیاپ لیک رذایت ٹس بیوں ےک] تحضرے“ لی ال علیۂ لم نے فا کیلیدامن زمعددہل ابا رابھائی ہے اس ل ےکر ہاڑکا 
انا کے پاپ کےاست پر دا واھل(یاری؟“م) 

اس حدربیٹ مل جو چند نام ذکرہوئے ہیں رپ ان کے یار دی با ینا ض درگیٰ سی اکرتورت وا یک جآ سائی ہو_ 
7 فرتعدابن الی دقاص کاتقی بعائی وا حطبت س وق ئل کی نے اسال مکی دوات سے ہبرہ وکیا اود آی نیل القدرر 
صعاپی ہد ۓگ رکف رک انرھصرے سے ندنل کا یہا لت کککفرکی حالت مل م یا اودحی * بد بت تھا او بی وہ بد تھا 

جرنے فزدداحد کے مو ررقت دوعال لی لٹ علی کیم کے داخان مرا می زم ۰ضرتسودہ کے پاپ 2 
اوران ز معہ کے بے نی حضرتسودہ کے نیقی برائی تحضر تسود یک رم لی علیہ ال مکی ز بیط مہ بی ۔اب' سدیشگ 
طرف؟ ےکہ نے ڑ مدکی لو تی سے فر اکا ک ےاج 2 پیر ہجوز مانہ جا لیت میں بد سو رقاکزالی ک: کی 
برولدرالز(ھرابی بر ) کانب ۶ سی زٹی سے خابت وت انس لئے نے اس ق مم نوستور کے مطاب ان لک کے کے نا دہ یل 
ٹئیکیاکہ پمیر ےادراپ ال جحفرت عو وصیم تک کت اس لڑ کےکواپ پیل میس نے ینا اورائ کی رو شک رناچنا نج 














([خادسہ _٠٢_ 6٥0‏ __ _ شود 
خ6 
ححفرتسددرنے من یک ہکےسال اپن بھا کی دصیت کے×طائن اٹ کا نویل یس نے لماادد یا خا نک الہ یہ !ٴ٠‏ 
ہے اج ز*حہ کے ٹل بد نے بی ڈوک یاکہم یمیا بالی ہےکیوک ہا اک ومہرت پاپ نے ایا لو نی تپ نوا مت 
دولوں کےدرمیا نآیک تناز کی صورت ہو گ۰ 

قرو دووں اس “الکو خحض رت لی ال رخلیے؟ میمت میں نےکر نآ تحض تال اذ لعای امم ےم جداین زہ 7 
ےنا کہ ہا دا پاٹ ہ ےکیوگمہ یر ساب را اعیا ہے ثابت :تا ہےادرۂاٹی ای ہےنھر راج ۔ یساب برای 
رف موب ہوتا ہے اورزانی کے لن حرد د۴٤ے)‏ 11 لی دضاحت اب الدس یا کی مین ل منرت الواما مکی ردایت 
کین ہ کی جاچی ہے _ا مل مین حعفرت سد کو تحضر لی ادن ماک لم کےا سم تم و اٹ نے سے پردءکیاک گرر) ۷۴ 
مل یتھا اک اگر چ ریلڑما شر ی٘م کےمطابقتہاربوالیٰ دا طو رکا کاب تہارے باپ (٣حت‏ ٹاجت بدکیابے 
اور ای ای کہ برق ےک یٹری محا لات می مشا بہت او رقف ق ران کا بارش نان دو کاچتں ک۰ شاپ یاددرھل ہے 
و یکیوجہ ےا سکاب کے خطضے بدا ایک مد ک یقت کےہطال بھی ہیاس ےا تاادرا۴ ۷ ابی ہے ک یتم ال 
کسائۓ اک 

ددسرکی ردایت کے خریالفادانے ولسد صلی فسراش ابیسے ال لے ہگ ددلٹرکاان کے پاپ کے اسر 
پہ یداہ دای درائصل عد یٹ کے رای یکا چا قول ہے می رادٹی نے ان الفاظ کے رلیہبردا' کیا تحضرت لی لعل زم 
نےعبداین زمعہ ےئن ٹس پیک مکہ دولڑکا را بھالی ہے اس لے سادرقبایاتھاکردوان کے باپ(ز٭حہ) کے اسر پ چھا 
داتھا) ان کے پستز یر پیا ہون کا مطلب پ ےکہاتتق را قر ایل اود بک دلادت کے زان می دولویڈئی ز ٣ح‏ دکی یت مل اورا 
ن کتضرف میتی نیزدولڑکاٹی کےگھ رب پیداہواتھا- 

عارقیدکاگورت کےساتدشادی کان 

تین تَرَڑج خابا ین اي قالیگاخ آایذ). هتَِك لزان رر ام کیم 

هی عَايل يَنه فَاليگاحٌ نال لال فِرَاشلمَوَلاھا عبت تب وَلیقا هن 

کر ا ََصَز الع ان لرَاشَْنِ لا اه غَْ مال عتی 

تی اود التقُي من عَيْرَِانِ لا بَُرُمَا مت يِوالْعنل. 
رر 

کرٹ (جگک کے جع تی عوقو میں ےکی عا رت کے ساتھشادگکرلیتا ےق یا فاسشا ہا 
کی( یل ) حا یت انب ے۔ا ریفس ای ول 5 سی درسفش کےساتوشاد کرد نے ادرووورت ال 
ہے تی لم 








' فیوضات رضویه (ملہم) 





شس ےعاللہ ہ2 ینکا جیا ال ہوا کیوکددہگورت اپتےآ کہ مبسڑا۔ یہاں ت ککرائ فورت نے انب ال ٠.‏ 
7 نے ابت ہوگا گت یچ وگدے کے اور اکر ال زا کودرست تر اررے دیا ا تاس صورت می دوغستر و ںکو اکٹ اکرنا 
لازمآ ۓےگا۔ت مال ینس ہی یہا ںت کک رہن لعان کے اغیر ہے ضس بکیأ کرک ہے۔ لا یا وقنتک . 
میس ہوگاج بک ککمل اس کے ساتشائل ہو ۱ 
شوت ضس ن ےتیل اتی ضر جات ۱ 

علامہابکن ف امہ حم رانڈدتھال یکاقول ہے لا رکرا ما جا سک راگ پم رد کے بس پر پیا ہواورکودوم شس ا ںکاگول 
کر ےق ہچ ےکیفبست ڈو کرنے دا ےکی طر می نکی جاٹ ےکی یکن 1ر پچ رت کے علاد+( نماد کے لشیر) پیداہوقاں 
می اتلاف ہے ۔اگرثورت بیو نہہواورزناسے پہ پدا ہو جا اورزالٰ ا ںکاؤگو یکر ےت کیا اس چےکی اض ہد تا کی طرف 
گی جار گیا ؟جمہورعلا گرا مکاکرنا ہےکسائی حالت مس بک نبت ا لکاط رف کیا جا ےگا لن اوران می بن ادگردہء 


ا می ءاسحاق ملین بن پیا دہ مالش تو ہک پچ ام( زان کی رف موب وگا) 


اوران امہ رم اڈ تھالی نے ااوعفیفہ رح اتال یکاقو لف لکیاے( مان امم نے الوضیفہرحم ال تھا ے رادمت 


7 کیا ےا نکاول ےج زمر شال مج اس بات ش سکوئی تر نمی کہ ج بکوقی مر یاعورت سے ز یکر اوراسل سے وہ 


حاللہبداوردوا تل بی هی اس سے شاد کر نے اوداس پر پردہڈا لے ر کے اوردہ برا ی)کا+وگا) -(ااخی) 9 187 ٤‏ 
نے بہافقیارکیا ہےک ہاگ کی مردنے اپ (نا کی ےکی ہت اٹ یکرن ےکا مطالبہکیا اوردہکدرت ال لک یدک ضہ ہو اس ہچ کے 


لاق ا سک طر فک دیاجاےگ-۔(افریغ(6 6857 ) 


زاٹی کے ےکی یت صاحب فرائ لکاطرف ہے اما 

علامہابن ق امہ رحمہ ال تھالی عنہکاقول سے :( پور کےقول کے مطابی اک رگورت زان کی بیدکی ضوع اس کے ےکا 
لاق زالی ےی ہوگا این ان سی بین ہم تھا کاقولی ہے جب ڈگ کر نے وا ےکوعددگا دیاجائے نب ا ےی 
ہوک ایروارٹ بھی ہوگا۔اورابراھیم رم انڈرتھالی ع کچ ہیں :جب اسے عدلگادکی جائے اوریائچردوذل کیا جانے وال گور تکا 
الک بن جا ذ ےک یضہدت ا کی طر فکردی جا ۓگ ءاوراسعاقی رمث تال عکاقول ہے :ال الا قیکردیا جا ۓےگا۔ 
اوزاہ یر عردوہازسلمان بن پیا اتی ےکی بقل ول ے) ِ 

اوداسی رع اگرثورت الک ہیی ضہ+ذا لکیچےکی انی کی طرفض بد تکرنے یا عم کے دوقول یں او یلیڈ 
علق مکافربان ہے :2 پچہناوندکا اد زان کے لے پرہیں) : 

ایال کہ خییلی ال علیہ نے ما اب رئش می جس سک وی ہے ا کا ار اردیاے کا کا واوراگرور سیک 











فیوضات رضویه (ملم) 
یوک نہ ون عد یٹ اے بیا نی لک لیٰ- 

اور رر“ شی تھی عنرنے احلیت مس پداہونے وا لپ ںکوان کے بای ںی شرف دیا مسج بک یاقاءاودرال مقام پر 
رس سن دای لک موق نیس .(اقتادیاکبری( ٥‏ ء 178) 

جم برعلا ءکرام نے ز نا سے پیداشدہ چک نت زالیٴ کی رف تکرنے می مندرجہذ یی طد یٹ سے اعتدلا لکیاے : 
عمرد ہن شعیب اپنے باپ د٭ اپ داداسے جیا نکر ت ہی ںکردسو لم کی الف علیہ لم نے ىرفیعفر ا کہ : بلاشب ظیااڑی 
یڈ ے ہوا لکیکگیسٹنئی او چی1 زازگورت سے ہوشئ سے انی نے ز اکیا لا اکا الیاقی :ال ےکن سکیاجا ۓە 
اورتی دو لکاوارٹ ہوگااوراگرو وٹ کاو کرد پاہے وصرف ا ںکاوگوگی بی ہے اوردو ود نی ہے پا ہے د1 زازگو رت 
سے ہو یا کچلرلونڈ کی سے )۔(منداصعحد من( 7002) مان مارعد یٹم( 2746 ) 

جحبور کے نرح بکی دی یہ ہے ۔ک بکرم کی ال علیہ یلم نے ہفیص لف ایا کون لی ےنیس اویل 
کادارث بن ےگا چا ایا لکانوئیچھ کرتار ہے۔اوراس میس شک نی کہ کی ھن کی طرف ضو بکرم یئم 
اوربڑامحالمہ ہے یں کے بادہ شش بہت سے احکاممعرتب ہو تے ہیں ملا وراخت :گزیز دا ارب اوراال کے نیعم وخیروں 
برعال اس بن ٹکالب لباب بی ہ ےک نا سے پیداشدہ چچے ےتا کی طرف نکر ن ےکاخ یی جمہو ملا :کرام کےموا فی ہے 
لھا ہھ برعلا وکرام کےقول کے مطابق ذف سے چداشدہ پچ ہے دولڑکاہ الکی زان کی طرف مضسو بن لکیا جا ۓگااورزی 
و سات مس مد تو سی سے 
ہوگا۔ 
ا دو نےکصسرتش۸افتدرظذہگم 

اک باندکیا ےآ تانے جیا مع تک اور ےت لکشم ریا یھ ھن ف5 
ایانس نے مردپےکوجن قزد ہآ کا کے اتال کے بعدآ زاد ہوا ۓگ اور پآ تا کاچ شجارکیا جا ےگااوداکہ پچیزندور ہاو اپے 
دالدکا واٹ بوگاء اب ما لک تقو حر یکوفر وش تکرسکنا ہے اور نہ ہبہ خلطفاۓ ارہ کے عہھ یٹ بھی اس پہ ہش تک وت 
تھا؛ چنا نہ رت ای ن۔عمربنی اودرخفرماتے ہیں :اع ات ولدک ئن سک جا ےگ ؛نراھی فردض تکیا اف ےگا اورن ہ کیا 
جا گا ادرنروراشت می پا جات ۓگا-آ اج بکک زند در ے ام ول ےت اکمتار اود جب مرجا ےلوہ زادرے_۔ 

انگ سے اس کے پیےیی ال ککرن ےکی ممازم تک کی ہے ایک حدبیٹ می رما کیا ہے : ما اہورای کے بے کے 
دزمیان جدائ یراگ قیاصت کے دن انشدائل کے اورال کےوب کے ورمیان جدائ ڈال و د ےگا ۔ کیااک ا نے ٥‏ 
اعت کر تے ہراس خوف ےعز لکر لیت ےک گرا ےم لک رکیاادراس سے بی پیدا گیا تو ہآ وع - 
کر ےکواہ کے رسو لگ نے پینزی خر مایا کیو ںک راس سےا لئفاع یآ زادیی ساب وت ہے۔ 












[ فیوضات رضویه (ہلشم) 
(وطامام مالک :تاب الععقہمنداحری کہ ۔ اع ات ری کتاب السی ر) 
: ام ول هد ن ےکاصسورت می جو تن بکایان 

(1) اتل اہول نے ہہ بات جیا نکی ہے :اگ کور تکوداراٹھرب ےگ رفآ کہ کے لا یا جاے اورد عابل+واد ي-رك٠لی‏ 
شس اس کے سا تلکاح کر ےکا فاسد زگ یونکہرال نورتہکاصمل اپنے 7 لاشو ہر سے خابت نب ہوگا اورخا تنب 
ج لی صورت یش اصول بے گرم بسک کی حافت می کو کورت کے جیا رتا دہ لک ادہ9 چاتا 
ے۔ 

زی مصنف نے یہاں دو الہ می بیا نکیاے :ہر اتی مر رک اع کرت ےا دہع مدباق 
لابا گر شس للا ولک شاداسی اور ےکر جا از ابی کر گے کہ فا اٹل ہدگا۔ ال لکا وج یرے :ام 
ولاداپےآ اگ فرش ہے۔اورا لکل اپآ قا ایت نے ۔ بجی وعہ ہے :آ قادوئی شی یکر ۓقذاس ہچےکانسب ا 1آ رقا 
سے نابت ہوگا ساب کرای ام ول ج آ7 ای خراش سےا س کا ا ماود ےکرد ا جاے قرو دا وہر ھی فرش من 
جائۓگی۔ا صورت می دوفراشو ںکواکٹ اکنل م1 نےےاا ورای کرجا یل اس لے یفکاع درس نل ہوگا- یہاں 
ایک ا تر اخ کیا جاسکتا ہے :دو ےکہام ولآ ا کی فرش قزارد گیا سے رو٤‏ عاطہ تال کے نیا حکودرست ت رائیس دی گیا 
جب د٤عا‏ لی ہوگی قو اس وقت بھی ا لکا نا درس تنیڑل بونا چا ۔ عا لاک ہآ پیبھی اس بات کے انل می ںک ہاگ رام ولد 
حالطہ نہ ال کی دومزے کے ساتحشا دب یکرنا جات ہے 

مصنف نے اس کے جواب میں ہہ بات بیا نکی ہے :اس صورت شل ام ول رآ قا ای فراشت ہوگی لیکن یفراش عحکمیں 
یی وجرے: اگ ر1 قاچئے کن بکیات یکر د ا یلان کے اقب راس ےکا نسب ا لآ تا ے تفع و جا ےگا عا لاک 
فرش عم ہو ےکن سکیصورت ملعا لام ہوا سے بجی وہ ہے:یہاں فراش م کڈٹی ہے تاس لے اس فراش کو" 
ریت رپ کے لئے لکشم قراردیا جا ےگا اگرام ولدجا ہو چائی ےا لکافراش لام ہوا اوسی دو ر ےم ا کا 
اح درس تننیں ہوا جرد ول 3ک خا لد ا ارہ ک کا صرکی بیز شدیارنا اھ 
ہوگا۔ 

علا مع لن تٹی علی ال رح ہککجت ہیں- ٠‏ 

عورتکا تام اب ت الب ہے اس ےا نس ہھکتا 0-7 دللدعا کا اح دوسرے سےگردیا دہ 
ہو اویل تنا جا ءوگیا جس اندیے ڈ کر قا کا یہ ےکردہ گا گرم لک پراتراواجب ہین جپ 
اک ڈیا کرت چا ےا وی تچوڑدے بیہاں ت ککہآ ےی کت ش1 جاۓ بد نیش نیا ںک ردےاودیشھ کے کے زم اسب ریس ؛پذا 
گراتبراے پیش ہرنے ڈ کر لو جا گر چا ےادرا :لک : بنا جا تا ےو اس رات مب ہے واج بی ۔زامیے 














فیوضات رضویه (مم) ٛ4۸ تشریحات حدليه 
حا حکیانذ اتب رای حاج فیس ہے ۔(درقارہکتاب الگا ) ۱ 
شموتلسب می زالی سے عدہ ا شاب مںتاعروظیہ ‫۱ 
ای طرم جو تنب کے محالمہ میں نیہ نےلمکن ہدنک اعقیاطاودڈ کی رف ا ماب سے چان ےکی لوشل اے 
اع اہوزیدد وی رم ا ےت کھاے: 

"'لَصْلُ عَِسْدنًا ان الويْرَةفِیْ ارت التب یع الْمرَاشِ وك ون الج مِنْ الہ 

لَا ہکن باْزّطي" .(تاسیس الظش 

جلارے یہاں اص بی کو تنب کے لے ( فلا کے ذریی) فرش کا ہو اوشھ ہکا کال ہدن کاٹ ےی 
الوا وی پرقادرہوا ضردرایں ے۔ 

چنال وقت اع ےلیک چا دا دت ہو بھی لن کے یہاں نب ثابت ہوا ےگا( شائی فل ل وت اضب: 
۸) اس رع زیشین مم مشرق دمخر بک فرق ہداود بظاہرذ دش نکی ملاقات ثابت نہ ہداس کے باوج دنب طابت ہو جا ۓگا؛ 
ایی ملا نکی طر ٹل زناکینبت سے بچاچا کے٠‏ ھی مسلمان پکفرکا نویلا جانے اوددائرداسلام سے نار کت 
جانے ےس امامابوعفیفہ رح الک درجنتاط تھ؛ 

ا کاندازوعلامسائ نأ مرک وحمالل نے دق میا نکیا لے ہف لیا جاسکناے ءا نیم ال نے کھاے 
کرام صاح بے اک ای اٹ کے بارے ہس پوچھاگیا ہتاھک ھی جن تک امیڈنیش چم کا اندیس ہ خداے ڈرن 
ٹیس ہوں :رات اور روغ ذحبد ہ کے بغی از پٹ ھ لیا ہوں اورا یی نکی شہادت دی ہوں جھے د یھ یں ق نکراپنر 


ہوں اورفترگزپپٹدرتاہوںء 
امام صاحب رح ہا نے الن تام باقو ںک تۃجیطربائ :فیا اک نت کامید داد ہونےکامطلب ی فا اکیرضاکا 





امیددارہوں ادرشئم سے :رڈ رن کا مطلب ہہ ہ ےکمصرف الشتحالی ے ڈرتا ہوں:اشتعالّی ے' ڈدن کا عطاب یر ےک خدا 


لمکا خط :سض رکوخ بد دادرت رات نماز سے مراونماز جناڑہ ہےہ بن کم یگوای تو حیدک گی ہن ۔ححفض 
رک ہے مرا مو تکونالپن رک نا ہ ےک مو تبھی سب سے بک تقیقت ہے فقرےیحبت کے می اولا دے مت ہے کیک کہ 
اولا تر آن میس تق راردیگیا ہے ؟ چنا خی اتضارکر نے والاککٹر ہوا ء ایام ابوحفیفہ رح الیل ہکی جن فراص تکو پوس دیا ا رن کیا 


کک پطھر نیم ہیں (الاخاءن دی :) خورکیاجا ےکی طر ایک سلما نکی طر فکفرک فی تکرنے سے پچایاگیا:ابھ - 


: اکرقال خودد یکغکااعترافکر نےتو پچ ی جار ملک ضرورت یبا یرہ جائی۔ 









آے ضاترط 5 
[ فیں ات رضویه (جلاٹم) 


مولوم کئیٹرکی شا دی اور کےا ا کر نے ک 2 


َال ل طرََ رَطی جَارِكة لم رَزَجَھَا جاز لیگاغ) نَا لیس یفراش لِمَولَاهَا 7 

کز ما ث ری لئے تَحب ین تر تفْرول اق عللر اذ تنعل بوتة نلِمَالہء 
ا جماز الگا قزر ج نب اھ بل ضار4 حِنذ اي عَة زا بُزسْت 
رَمَهُمَا الله ۔وَفَالَ مُعَتَد رَۓۂ الله ا اجب لٌے ا با عتی یَسْيِِنَهَِانَه 
اخْتَمَلالفعْل بمَاءِ الَولٰي فوَجَبَ التَزّه كمَا فی اليرَاء .وَلَهَُا او الٰ موا 
2 و می عو ات پخخلافِ اليْرَاِاَنَه 
ڑم علق 


۱ 5 :اور ٹس اپ یکیت کے ساتوحی تکرے او برا لک شاد کرد اح درست ہگ ۔کیوکہ یہاں پردہ اچ 
1 قاکی' ام ول “ایس ہوگ کیک اس صورت مل اکر دہ یٹلم تی ےا ال کاب دکڑے کے ای رفا تی ہوا" 
اتآ اپ بات مازم ےک ہراپ نل کی فا نت کے لے ا لکانترائکر نے جب بیفکاح جائنھہ رات شو بک یق حاصل 
ہوگااتتراء سے پیا کین کے رات کر نے۔ یما مالوخفیفہاودامامابولیسف کے ز دک ہے 

اما رف مات ہیں :ایی مرد کے لئے یش یہ بات پینڈنی کرو ںا ایگورت کے اتھکر نے جب تک دو کا 
برای سکر اتا ینک اس بات کااھال موجودہ ےک دواپے آ7 کے نے کےا تیم شخول ہو(لچنی علیہ ہدچگی ہو قا کا٠‏ 
پک ہواامیط رع لازم ہوگاجط رخ با ن ےکیصورت ٹل ہوتاہے بالن دفو لاس نین تفرا کی دیل یہ ہے :میا 
کے جوا زم فا رون ےکی نشالی نے ۔ اتا امیس دا جا ےگا نی اباب کےطود اور نہقیادجوب کے وریہ 
خ یر کا ماس کے برخلاف ہے کیل و ی3 یدص رے کے خھل کے رای بھی جائدے۔ 
شر لات اسل می کے مطااق امتبراۓ رانیم ھن : 

ش ریت می اقبرا کا مطلب ہےلوڈنی کے ڑگ رکیل ے پا لس کٰ اق ہیکرش 
کیککلیت می سکوئی لیڑ ی1 نے خواوا نے ا کور یداہ ائسی یت می کی ہوء ایا نے ہک ہواود یا مر اٹ مکی ہوقای ‏ 
شأصسکواساویڈڑی سے اس وق تک جحا گرا یامسا گر ناد ہاو ہلیناوٹیرہترام ہے ج بت کک رتجرا نکر لےجنی اس کے 
نٹ1 نے کے بعدای شی جاۓ گرا کی1 اہو یا تن ےکیصودت مس اس پر ایک ہدک مت تگزرجاۓ اوریا 
















فیوضات رضویه (مرغ) 
حامہہون ےکیصسورت مل ولادت نہوچاۓ- 
اور استبراءپ ال ش کر ضروری ہے خواوود کروی" و بویا گور ت ۓے کیو نی ابا میرم پا 
تابان بر کے مال سے ہذ رب ورالفت وی روکیوں جال ہو ہوا گر چان صوتقوں نٹ تک کا تقاضا تق ےکر تجراوواجنب ۔ 
7 بونا چا ہے .کیہ اتبراء و شحست نے کال طریقہ سے ا کے د کا خی ر کے نلغ سے پاک دنامعلوم ہو چان اک را 
کےنل ای مر کے نطفہ کے سا تجاشنگا نہ ہداو راہ ہےک۔الن صورتقں شی خی کے لف کوک اضالیئیس لیکن چو ے 
صرح نس ےک ی1 تحضر تل ارڈ علیہ یلم نے اوطاس کے نزدہ کے موع پر حاصل ہو نوالی لوط یں کے بارے میں فبا اکر 
خجردار ھا بمراون کی سے ال وف تک محبت شکیا جائے جج بکہاکئ کے ولا دت ضہہواجائے اور رعاللہ سے ال وق تک گ بت نز 
کی جائے جب ت کک را لکویک یف ہآ جائے اور ا ہر ےگا لوڈ یوں میں پاکروبھی ہو گی اوراییلون یا بھی ہو ںگی جو 
پک وکی لف ہ کے اختکا ط کا شا یں مر سا یھ واج تراریا 
ہے۔ 
شر ےئ و کین 

رہ یاونڈک از اککرنےککوکخوی خر ےو کپ د نے ہس کت تکرے۔ 

اورسفرییش نے چان ےکا کرای لی ےآ یا تحضر یل لعل کم نے حطر من شی اذرم کو وشردن ما ریت عایڈی 
گے کیں نمی اپ ساتھرکھاے ۱ 

آ ےردایت میں سدالروجامکا ذ٦آ‏ اس جوھ ید کتبا ایک مقام تھا یح سکاذک رآ یاہےء جوولی بیس تا رکیاگیاتھا- 
ہیی ود ویر ماک نایا جا ا ہے باب کے خر می جحفرت امام فارگ تم علیہ نے سور مویو نکی ایک7 یت ک۷ا 
نی کیااورا کے اطلاقی سے نیا کہ یوون اورلویڈریوں ہے مطلقا جا ربت حرف جھائاشبرارسے پل 7ک 
حدی ٹ اد ےا جات ددم ہے“ کی ہت ر وت یں کرد :- 

اورما مین بصرکی رم راہ علیہ ن ےکا اکران یی کول حر بی سکاڑسی با حدی یکا( ان سکان الگ ) سم 
سے اگ اوران شی الما ےبھ۰اکہ جب انی باندی ج سے ول کی جا چا ےہ ہکا جائے بانچ جا یا آٹادی' 
جائے و رای یف کک ا کاچتبراء کا چا .باورکنواری کے یےامقبرا مکی طرددتت نیل ہے عظا ون ےکہاک اپ حا ل‫ 
با مدکی ےش زمنگاد کے سواباتی آشم ےنا ند حا لگیا جاسکتاے۔اشتاٹ نے سودومومنون می فرمایا گ اپ ول سے یا 
پانخدلیںنے۔حدمفلر2238 ٦‏ : 

سد وس سس ارات ہار 
ےوران بن ا الیک نشی ان عنہنے بیا نکیاککہ جب زکرم سی لعل لم شرف لےاورا ھا ےک 





ا ئنۓ 





[ فیرضات رضویه (بلا) 
کراد با آپ کے ساٹ ےم فیہ بت یی بن اخطب بن التب کے نکاتتری کک ۔ا کاو برفل ‏ وکیا تھا۔ دوشود ای 
یں رسول ایی لعل یلم نے میں اپنے لیے پہندکرلیا ۔ پچ ررواگی موی ۔ج بآ پسدالردماء پل پڑاہوا- 
اور پ نے و یں ان کےسراتوخلو کی یراک چھونے دترخوان یس ارک رکرو اوررسول ایی اع ںیلم نے 
عحا ہر ےنرم کراپ قرجب کے لوکو ںکوولی کی خبرکر دو عمنی شی الش ینپا کے سات تام مکایچی ولیمہرسول انڈیصی اولعلی لم 
ن ےکی تھا۔ پر جب ہمد نکی رف ہت نے د یھ اکہرسول انڈیسلی ا علیہ یلم نے عباء سے عفیشی انڈرخنہا کے لیے 
۱ 4 
رت نی تی یبای اخط بک فی ہیں ۔ ےکنان یش نہک بیدیاشیل اور کزان ددی یہودیی ہش نے بہت 
ےےخزانے ز میڈ لن ڈ کرد کے تھے ن اود یہر کے وقہ ران س بکوپ شید وکنا تھا میگ رآ خحض یل الف علیہ بل مکو تی 
لی سےاطلا ما لئ ۔اورکن تےکوخوداہی کےقو سم کےاصرارپ کرد گیا ۔کیو ںک اکنخربائے یہوداس س ابی دک ترکتول سے 
زالاں تھے.۔اورآ رج شکل انکور یموق ملا تھا می یا کنانے پیل ایک خذاب د یھ تھ اکب ندرمر یکودش ہے جب 
ہو نے پخواب اش کناز سے یا نکیا کی رکانرنے یکر نیدلا سلا کا ید گان ےس ہہ 
ایک زددکا نچ اراخب رن اق ای تبون میتی او رات دجن یی سے ح نیتم لاد کی ن: -_ 
بع ریس7 تحضر لی ال علیہ 1لوا نک را اتی معلوم ہو رت ار الام کے نائد نے تن ۃآپ 
نے منرت دح یی دشیی ال کان کے مات لام دز ےکگران کے دای نے1 ادف مادیا۔اورتوزاۂ نے 
خوا بکی نا ء بآ پ سے شرف ز وجیتکا سوا لکیا 7 تحضری لی اف علی یلم نے اپنے رہہ م مس انکوداق ل زایا اوران 


لم بھی ا نکی شرافت کے یٹ انا نکوزت ناس عطافر ای اس سفرقی یس1 پم٥لی‏ علیہ یلم نے ابی یا ارک سے 
ان کایردہکرایاادراپے اوف کے پا جیلےکرا اٹہ بماد یا ٹس بحفرت فی شی ال گت ہانے اپنا پا ئل درکھاادورلونٹ پر سوارہد 
یں .50ح یس انہوں نے وفات اک اورجنت ا اق می ردنا ککاگگ۔ 
حفرت امام بارگی رم ایی نے نے اس حدیٹ سے بہت سے مسا لکااجخ ان فرماتے ہو ےکئی مگ ا ےم راو ر موی 
نخلف یاے۔ یہاںآ پ کے بش دہ یلا یجنک نک ذک رپ نے تر جم لباب یل ف ایا ہے اورووسب ا عد یٹ 
2 سے وت بت ہوتے ہی ںکرتض رت ضس شی الع نبا لوڈ کی یت مآ تیں پ نے اف کو زاوفراااو دسر“ ماپ 
ن جمرا:رکھا.اجی ے ہا کا محمد تابت وا : 
علامہعااوالد بی تن علی ال رح کت ہیں- 





بردہکرایا۔اوراپے اون کو پا یٹاک رانا نہ چا دا نشی الع نپا ناپ نو ںآ مل ال علی بیلم کے مخ پرزکوکرسوارہو ‏ 


کامبرا نآ زار دا ضر ت می شی لڈنیہ عیدفدارا یکم دوست ایت موی تحضر نلیا لی ۱ 










[ فیوضات رضویه (لام) ۱ 
جس بای سے وگ یکرت تھا ا سک جیا ںی س ےکر دیا شیا ہوگیانگ مالک پر متبراواجب ہے ڑا جب ال کا نکا کر 
انز ڑگ پچھرژدے بات گے ایک تش1 جائے بونج نیا حکردےادرشھ پ کے ذم انی ؛لپااگرمترے : 
پش ہرنے وک ل2 جا یرنہ چا بے اوراگ ا لگ ینا چا تا از اقب راصس٢خب‏ ہے واج ماس سزامی ےئا نکیا دتبرا 
کی حاج تی ۔(درتارہکتاب الاج) ۱ ۱ . 
لو یں کےس ات اصتراء کے بخیر جا کمرن ےک یکم نحت 
حرب یش دشار یقہ جار تھاکہ جولونڈیا ںگرفارہوک رآ خحِل.ان ےر جائ ھت 
تھے اورال لی عامہ دظیرہعا ل کلت یں کرت تھے رسول اوڈپڈپٹٹھنے ا سط یکو الیل ن جا قراردیااوران لوب ہیں 
کومطاۃعورتں کےیعم یش شا لکرلیا شیج بتک خی رما لوط لوں برعدت جیٹس شیگذد جاے ادرحا ویڈیو ںکا مل و 
بوجائۓ ان سے ای مکافائدواٹھانا چائزنی ہسکتا ہا کرام خزدات بی ال یگ مکی شدت کے ساتھ پاین دک کرت ت :ایک 
ارت روش بن طایت الصار نے مخرب کے ای کگاوں پرتملہکیامال یت کا کاو قت کیا توفو نک بدا تفر ال 
من اصاب من ھذا السبی فلایطوء ھا حتی تحیض ۱ 
بیلوٹڈ یاں جن لوگوں کے نے میں٦‏ یی جک انا نآ جاۓ ددا نے ا ری دی دش سے 
ککمانیں نے فرمایا۔ ٠‏ 
سی وو و ان الله صلی الله عليه و سلم یقول قام 
فیٹا یوم حنین فقال لا یحل لامرء یؤمن بالله والیز م الآخر ان یسقی ماءہ زرع غیرہ 
یعنی آتیان الحبلی من السہایا وآن یصیب امراة لیا من السنق خنی یستبرٹھا _ 
(ستراینتبل) 
لوا ںغم سے دی با تکتا یں وی تے خودرسول ایی ان علیہ ۳م سے ےکا ہ ےآ پان تن کے دن فا پل 
اود قیاصت کے دن پرانمان لیا اس کے لے می چا میا ںکردومر۔ ےکیکصیی میں7 ہبپاکا یکر ے مین عالمدادرشرانڑوں ے 
غزرطرار ق مارارے۔ ٰ 
نی انرام کے ہما گر نے بروقیدکایان 
ححفرت ابددردا کت ہی ںک ایک دن ٹہ یکر صلی او علیہ م ای جورنت کےقریب ےک در ےجس کے لی ولارت 
جو دالیآ پ لی ال علی لم نے اس کے بارے می دد اف ت فر با کہ ولآ ازثورت ہے پالونڈکی ہے ھا نے مت لکیا 
کیخارنخ کلیڑی ے؟ پنلی سے می ہکا نے عون کیاکہ ا ںآ پل 


لیے 








فیوضات رضویه (مِلام) 
علیہ رکم نے فربایائش نے اداد وکاکی اٹ برای یلحن کروں جواس کے ئقی رم بھی جاۓ نی یلت جو بیشہ 


رہے ایی ودک ا کاٹ کی کے مرنے کے بعد جاتی رہ ذ وک ط رخ اپنے بے سے نمدمتکو گاج بکر بی سے فلت ۱ 


کے ےکنا ا ںکولام بنا نا علا لیس ہے پااسکو ںط رر انا ار قراردےگاج بک تیر کے بی ےکواپناوارٹ نان عطا ئل 


بے( مل ریو شریف:جلن:عدیٹلبر 531) 


تحضر تیل اش علیہ ےئ امن کارا یں لوف را اک تب ا نے یڈ سے مہات 
تل میں ا سکیحکیت می سآ کی تاس ات راءکوتر ککیا حا لاک دوڈٹش سے دس ظ رر اپ نے سے خدم تک کا7 ڑپ 
صلی اوشعلی ا لم نے ا ارشادکے ذریی نک اجبرا اعت کےس بک طرف اشارہق ریا ےک کاعال بی ےجب 
کو ٹس انی لوٹ سے اف اقبراء کےعحب تکرےگااد رای سے پچ بیدا ہوگاقذاس پچ کے بارے می یاباال ہوگاکردہ 
اہن ےنلڑے' جس سکی لیت ےگ لکر یی پغی متام کے_حب تک ٹیواٹ ےکیکلکیت لآ گی ہاذ ود ال صورت ٹش 
موی س کیج نے بہراستراء کے ا موی سے جماع اکیاےاس بے کےنس بکاآقرا رکر ےگا مکی مہ ک اک پچ میراے 
تپ کتقیقت ت میں دہاش کے طف ے؟ یس ہو1 ہاں سک وا ابا ط ربا ایک دوسر۔ جج سے پکااپاوارٹ 
بنانالاز مآ ےگا جوترام ہے اورائس پر وواعنتکا تن دیدرت ہوگ کردا بی نب ے١‏ انگارکرد گاج بک دا 


ال کےا تی لت می دو برا کا ٹا ادا ار انی بے سے خلا یکرانادرا چان نف کرت لالم ےگااود ‏ 


7 بھیاح تکوش نکر نوا یصورت ہیےلہذ اثابت وا کٹخ حال کے لے امقبرا رایت ضر در ہےے- 


زاہیگورٹ کے سا تحدشادیی کا ۴ 


وکنا رڈ ری اش رَكة بی َمَرَرجَھا لہ اَوباھا قب او ِسَرَِيا تفم ء 
ھ٣‏ ےم 


وَقَالَ محمد شس و رت 
زمر 


ب٘یطرئ !کو سی ور تکوذ اکر نے ہوئۓ دیھاو برا ئورت کے اتاد یکر لےقوا مرد کے لئ 


: بات چان ےکر ا کورت کے اتبراء سے پا کے ساتھ و کر نے بین دفو لا ت(لام الوطیزادراامالویسف) 
: .ینز دک اما مجرفرماتے ہیں: :یی می بات لپن سکرتاکااک مر سم جروس 


ون کا اتب رای سک رلیتا۔ ا کامغپوم ددی ہے جم پیک ذکرکر پچ ہیں۔ 


۱ تن یش کےسقبراء تٹأئل ؤ مرن کاملنا 


تر کچ یں ١‏ :اواگرحوزت مرڑےڑنا اککڑےۓء پا نکا خاوندزنا اکر ےن عاممائل پمستول کےمطالنق 


6۴ 





[ فیو ضات رضویه (یر) _ 
میا نیس ہڑگا ال لع ان و 22 مرج 
بیو یککھوز سب تراردیاے۔ 

ان کاکہنا یئ میرم رائۓے کے مطااقی ال طرن کی ور تگورک نیس چایے ؛کیوکہ خدشہ ےک دو ان لکا بس خر 7 
کرچی ادا شی ولا ےگ نک رگ دو کا .--' 

ان من ررمرائڈ کے ہیں : تلناہ ےننس نے اکور تکدن نکاس ؛ تر ام ہون ےکی وجہ ےکی بلک دد ہے لام 

اخ کے انس کی ای مگ : 

اىاماج رحاش کاقول ہے :و تج ن نر ل سےا لکاتبراء رق سیےلشی راس سے پشتی اور جمائع نکر ین ایت بی ےک 
ایک یخس کےہ اج سی ا سکاب رام رق مکانی تب'.( انف امن تام( ۸9 .( ۰585) 

اورتشاف التی یش (ر نے " ورک نول کل یا ارت کر ےت فا لف نیس ہوتا یا اک رد انی کے 
رخ لکرنے ےا پا مو زاس اتا نین وگ ءا ور نہکی انل کے کا شس د ہنا رام ہوتا سے پیض نہیں 
نے رام کے اع ہماع تک کہا ا انہوں نے ال ک ام مس جیشہز ابی فر نکر تے ہو ئے ایا اکباے 

ول والوں نےعمروین اط یی شی شی ع نکی در ذ لی حدبیث نے استدلا لکیاے :وہ انت ہیدہ 
گی ااوراج۔ سپ وھ ہو پا رسو لکرممسلی ائقہ می یلم نے انشدک یت دنابیا نکی اور وع بح تفر مات ون ےگہا: 
گور ں کے ماھداھاویہتزسلو کیا اکر ہکیوکنزو تار ے بات نت اورقیرئی ہیں بت انی تکلیف د سے کے ما لنٹ ؛الا یکر 
اگروووڑ شک سمکریی ود کی رک : ول تو ان کے پا مت چازواوراستر میں انی مر چوڑ دوہاو ری ماروکان ور 
زم ےار ڑکج ڑے ا راگرو ای ات ما لی و ان کے خلا فکوئی را ش می کرو ۷ 

علا شی عون احویں راتا عدکی ا حدیٹ ک ےیل کچھ ہیں اسے ان ماجراو رت مھکیانے ردام تگیااور 








ا ےپ اہ ے :ادا تال لا تباب !یوبن ال کے الات زنرگی کت ےکچ یں اوخ پتلق 
2 5 ,۲60,۰" 
۱ آزاروباً نی کے اختلافک اتقجرا کا مان 5 


یک سی لعل والہ لم نے خزود اوطائ می حاص لکردہ ایک لوظ ھی کے با ےمد نکاس سے اس وت کک 
ازددائی تعلقا ت قائم ند کے جا کی جب کک اتیک مر نیف آ نے ےا کا "اتب را 'طہجذ ہا (لشنی یلوم طہہو جا ےکرو+ 
عا میتی ے:) آاداورلون کی کے پارے میں اصراء یس فر قکیانکیاہے ۔آ زارماثز نگ“ برا وت نگل نیل ویروں ‏ 
سے تاس دہ پاک ہو جا اوزلوٹفیکاتجر ایک یگل نیش سے کی گی کے بدہوتا ےت 


ےل 








[ فیرضات رضریه (طلثٌم) 
ہے 





پپی تلق ایاصتکایان 
علامہائکن فلرام ہنی رص ا کے ہیں- خول کے بفی رم ینوں کےساتھولزت حاص٥‏ لمرنے می ںکوئی تر خ نہیں ؛ک 


۱ نت بد راد برک امت دارد سح اورووال م نل ہےءاوراس یب یک گند 1 کی اترام کیاگیا ہے اور ید( مڑ ِ_ 


پا غانکرنے دال مہ  )‏ کے ات خائ ہے :اس لیےقرمتکھی اس کے ساتھ نا ہوئی ۔(انف ان قرام( 77 228), 
اوداگاسائی راغ کیچ ہیں * :جا یا کےاعیام م کور تکوزندگی ‏ م ےلیک او ںکک دسجنااد چو شائل سے؛ 
کیوگددطماددجما تد نے اوچھونے ےجھی اوہ ہےءاس لے جماخ اور شی کی حلت د کاچ بدنے کے لے پالاولحلت 
مدکی( بدائی صاع( 2 ر .( 91د ) 
اورابکع عابد ین سے ہیں * :ابو لیسف نے اویغ سے دریاق تکیاً یاکک نٹ انی یو لکش رما کیو ۓ اور یو ی خاوند 
کی شرگاہکچھوے ت کہا مت پیدا ہو کال می کوئی تر ں؟انہول نے جواب دیا ٹیس اید ےکر مل 
تیج لگا_۔(رد المحتار (6 387(.7) ۱ 
قال ابو زکریا بن أبی إسحاق فی آخرین قالوا :تا أبو العباس الأصم انا الربیع بن 
سلیمان نا الشافعی :نا سفیان عن یحیی بن سعید ءعن سعید بن المسیب أنه قال 
فی قول اللەعز وجل :ر الزانی لا پنکح إلا زانیة أو مش رکة والزانیة ل ینگیچھا إلا__ 
زان أو مشرك وحرم ذلك علی المؤمنین ) ۔ إنھا منسوخة؛ نسخھا قول الله - 
ص ٴ179عز وجل : وآنکحوا الأیامی منکم ) ؛ فھی من أیامی المسلتین . “ 
قال الشافعی ز رحمه الله) فی غیر ھذہ الروایة :فھذا :کما قال ابن المسیب إِن 
شاء الله وعليه دلائل من القرآن والسنة : 
وذکر الشافعی ( رحمه الله ) سائر ماقیل فی هذہ ال‌یة وھو منقول فی ( المبسوط ) 
٭وفی کتاب :ز( المعرفة). 
ایح ہک ہار ےم ایاگ 
قال (ریگاخ اط لپ وَخَُرَآَنْ يَقُوْلَلامْرَاوِ يك کَذامُدةَِكذَ یر 


المَالِ َال ماك رَِمَۃ الله َ‫ :مر جَابز اه گا تما لَقٰی ال اَنيَکَرَ اي 


2 سے خر 


یت اشغ جم ع(۱) الصَحَاتة رَضِی الّة لی عَنَهَمَْْ بَا رَيیٗ الله 











ے2 حا 
َنهْمَا صَّ رُجْرُع لی لِم تَکَرَرَالِجْمَاغر۲)۔ 
تج 
فررایا:ادرزکاح "تال ہیے۔ااس سے مرا ادیٰہے :مر زودت سے ہ :نیش ات ے لی کیےئوس می اع ےمم 
ےک کرتارہو ںگا۔ امام ماک علیہ ال رح "مات ہیں :رہ جات ہے ۔اا لکی دیل یہ ہے :مہ پیل مباخ تھا ا کا یضورت عال 
اق ء کی یہاں ککرا لکزموغکرنے وا چا رہوجائۓ۔ ہم م کت ہیں:ا سکامنسوغ ہونا مھا برکرام کے اجار کے 
ذریے ثابت ہے۔ جہاں کک معقرت ان عراس ریش ادڈکن کال ہے وا نکابھی موا ہکرام ماشہ مو فی ککیاطرف رجو 
کرناباہت ۓےابزااما رامتررہ+وگیاے- . 

* اصرحہ مسلم نی ”صحبحه“ فی باب نکاح المتعةعن ابی نضرقۂ کنت عند جاہر فائاہ آت ففال: ان ابن عباس وابن الزبیر اعتلفا فی‎ )١( 
)٦( ۰۷/٢ الہتعتین نقال جابر فعنا ہما مع رسول الله هك ٹم نھاناعٹھماعمر'فلم نعد لھما' انظر 'نصب الرایة'' ۱۷۹/۳۔۱۷۷ و "الدرایة“‎ 
_ انصسرج الشرسڈی فی ''جامعہ“ برغم (١۱۱۳)عن ابن عباس رضی الله عنھما قال: انما کانت المتعة فی اول الاسلام' کان الرحل یقدم البلة'‎ 
لیس له بھسا مسرفۃ 'فیتزو ج المراۃ بقدر ماہری ائہیقیم' تحفظ له متاعہ' وتصلح له شینہ' حنی اذا نزلت الآیة (الا علی ازواجھم او ماملکت‎ 
ایىماھم) قال ابن عباس رضی الله عنھما: ''فکل فرج سواھما قھو حرام“ قال الجافظ ابن حجر فی "الدرایة” ولا یسح ھا عن ابن عباس فان‎ 
من روایۃموسی بن عقیة وھو ضعیف حدا لانه لم یفت بھا وقال: والله ما بھذا افثیت وما ھی الا کالمیتة مسا ولا تحل الا للمضطر انظر‎ 


٠۹/۲ دای“‎ 


اش کےنزر یک تد( بکار)کےاخام 

مروف شی ص فرح نمض ری ا ہکا خی یٹ لکعت ہیں- 

منلا ارت کےساجتکر کرابت حا لکرنے کے لئے ای تب کک ہے- 

منل قالط داب بی مرن جیورت سے کیا ہوا کے اح چمچ ےزید امت کہ در ےر 
یرد + ران ×جاۓ- 

سو فا ا گر تی پیٹرا رط حا کر ےکیٹو ہراس ےجواصعت شرکر ےق خظراور 
ا کی عامرکردو شع ہے اورشھ ہراس سے فقدوسری تی وا لکرسکت ہے بن نکروویحدس رای ہو جا رش ہراس سے 
یامع ت لگا ہےے۔ ۱ 

مت ۸د جس ورت کےساحدت گیا ہوخواودہ ای ہوجاےےتب بی خر ہی ەکا ینیقی ےنکر کہا نے 
عقد تہ پالسی دوسرے لان عقلی اس با تک ش رط کرد ہہ ایا رر ال وت خر یکا تار ہے جب لق جائز 
رش کی ہویش طییہ دوتقجائزباتی رسے۔ 





رر حا 
متل ۹ ۸جنک وت کے سساتدت کیاکی ہدوہ ہم استری یکا تس تی سے ادرشوہرے میراٹ پیل اک ہے ادشجر 
ای ے پ ران اناگ یلٹا ےک شر یئک مور مر چس نے ایا شرف نام ود یرٹ 
إ:ے۔ 
م۹۰ جیورت سے جک یاگیا دوگ چراسے بیمعلوم نہ وکد ٹر جاور ہم پست ری کات نیس رت اکا عق سے ادر 
یں وجہ ےک۔ودالن! وہ ×اے۔ 
منل۹۱۳ جم رثورت سے نہک یاگیا ‏ دوش ہرکی اجازت کے اف ےپور پیر ناک راس کے پاہ نین ےہر 
کا ضائق ہود ہا ہو ا کا یبنلا حرام ے_ 
م۹۲۴ اکرکوکی ود تکی مرووونل ہنا ےکن مرت او ین رق سو ا کا ٹوداہپیے ساتد دہ بڑ ےادردہمردال 
کاداگ عقد اپ اتپ لے یا معین مدت یامقررہ مر رکے لاہ یرعنقدعہ پڑددےت لے پاگرو رت ا لک ابازندے 
د ےا حق دم سے درت پا پل ْے۔ 
م۹۳۲ باپ اددئر ئن جائےک فرش ےلیکا مت زی رت کے لئے ضا ای ک گند کے لئے اپ امے 
سے مےکردبیں جولذت حا لکن ےک صلاحت راتا ہو یمترچً اود پاپ یا دادااسں بے کے دہ لح ت کا خیال رکچ 
ہدئے قد مد تگودت کپچ سکت ہیں ای ط رر باپ ادا دائر من جانے از ےس کا عق دا اری بے سے 
سیت ہیں جس سے انت ای ا ہا دو سو می رد کرٹ ھک مدے :انا چا 31 یں کول نتسان 
دینج 
میل۹2اگر باپ مادادا یلیکا تر بن جان ےکا اض یس ےگردیی جک ولک ددسرکی یپ وداوریعلیم ہو 
ووزندہ ہے ام ہا اگروولڑکی ختقدی حر تماقا ہوک راس سےلزت اٹھائی جات ظا برا حرم نا حاصل ہوجا گا 
پاں گر بددرٹش پعہ چ ےکزدولڑکی زخ ہنی جو عقدباشکل ہے اودو لک جومقدکی سے بنا تر کن نے ہے تاحھرم ہیں۔ 
مل ۹اگ رمردفیرداھی از ددارج ں برت رت کویشٹی راگ رای نے اس کے ساتیجیا مع تک ہوتذ اس کے لے ضروری 
ہک ددظام یی جن کا عیدرکیاتھااے دے دے اوداگر ای نے ا کےساطواممت نک نو ۃ ضرورق ہ ےکران چزہ وں گا 
آ دی ہدارا دےاورا اتب ہہ ہےلددعمام جس دےدے۔ 
منل۴ ۹ مر کے لئے جا ےک ہج قورت کےساحتاس نے پیل کیا ہوا قرکی رت تام ہوا ہدیا نے تخل 
دئی ڈنگن مد تک رت ائہی پورگ ضہہ وگ ہو ہا سے دائی عقرکر لے یاددبار وت یکر نے۔(ا ڑکا شی فا کےاخام) 
ثیائ حت کی حم ت کے د لاگ لکایان 
حر رت کر ادج کت ہی ںکردسو کر سیف علیہ مم نے تہ رکے دن کودخون کے رات مت کر نے ے“ فرمایاے 





[ فیوضات رضویه (بلاڈز) ( 
ر1 مرو سس یتوه سج 
ےعمرادوودرس ہیں جولوگیں کے پاس رج ے ہیں اود ہار برداگیاوظی رہ ک ےکا مآ تے ہیں ہش یھ ار سکوگورش کت ہیں علال 





ےا کاگوش تکھاا جاسکتا ہے( بفاری وسلم) موم شہریف: جلدسوم:حد یلم 383 
می متعیندت کے لے ایک تین رٹم کے کل نیا نکر ےکوت کے ہیں یی ےک تی کسی عورت کے ساتھ کرک رماع 

کر ےکہفلاں مرتمشلا دوسا لگک ات دہ یں ملا ایک پادروپے ) کے وش تم سے فا ند داھائ ںگا لان کایخا طری 7 
یی اسلام ‏ !را باہش چا ڑاگ یعدیشڈاہقرارہ دی نگا۔ 

لا کیجت ہی ںکہ مہ کےسللل ہم شتققی بات ىہ ےکتعہ دوم رت علال ق ار ی' گیا اور دومرجرترام ہواء چنا خےکہگی مر 
جک خیرے سی جہاد ہش جب تج ردگی و ےبخقت پان ہوئے یہاںک ک کی لوگیں نے رعو لک رسکی الفلیے 
لم ےت یکران کی اجازتطل بک ات آ پیل الف علیہ ؤملم نے ئن عتعہکرن ےکی اساذت دے دگی. چھر نک نہ کے ون 
جرے ہکا داتعہ ےآ پیسلی ال علیہ یلم نے پمیشہکے لے تن گوترا تار یاچنا خججواز کا ا ہو نج احادیٹ ےثابت ے۔ 

ابی سلسہلہ یس حضرت ابی ن گھمرنے انی روایت یش مہ ذک کیا ےک جھ سط رع حجالت اقطار ٹس بچھوک ےکومردارکھان ےکی 
اجازت ہے ای رح اسلام کے ابتائی ز انی ا رہش کے لے جوبسب بتجرٹنسی چا نکی وج سے عالت اضطرا کے اگیاہو 
میراجازتت یک رود ترگر نگ جب ریش پیش بی کے لئے بیترا قرارد گیا ) نچ رسھاہرنے ادا تیور پر یفیھگیاکہ 
دہ کےطور پر ہیی فا ہوااسے پا لق راردیاجاۓ- 

اس لئ پردور یں تام اب اسلا مکااس جات رجا داناقی رپا ےکہمتعبقرام ‏ ےکی جا برک یا فا ماورکیا مر شی ن بجی کے 
دک اہ کا تام ہون یک مق مہ ہے مھا ہی صرف این عیاب پپیے اضط را رکی حالت میں مت ہکومباح کن تےنگر جب 
حر تی لی نے ا کت تید یی اور کی داب حرمت سے ا نکوواق ٹکیا حضرت ان ھا نے ا تقو سے 
رج غکرلیااوردوٹھی ان کی حرمت کے قائل ہو گئ چنا طف تا نبا لکا بات( ےر جھ کنا حد یدنہ 
کیاکابوں میں کور ے۔ 

پرا یف ت۱ یک ایک شمپورت ین اود ادۓچے دج ک کاب ہے ءال سےمسف پاکل انل اونئی بت پکند نی کے 
افبادےفقباءکی جراخت میں سب سے بلندم رر حیقیت کے حا ل یکن :داہن ےکرح کے سلسلہ بی اہوں لے نت 
امام مال ککی طر نةل جانگ جو تکی ہے ووا نکی عضنیلی چوک ہے دمعلومانہوں نے ہہ باتکہاں دی کلام 
اک ہت کے جائزہونے کےقائل تھے .امام ماک بھی ضیکواسی ط رع حرا م کت ہیں ج سط رع تما ایل اسلام کا اس پہانتاقی ہے 
تارف این ہے ہد رین ڈکد ہما اك کک طرفقول جوافتکو کیا پگہ ال یکے طول ھی بی 
کنا ہیں حالیف ہ وی تقر ا بش اھ لوا نگ رنالا زم ممچھامیاے- 














٦ 


۰ چٹ 
حطرتہببرد ری اللہ عنہ ےرہ دایت سے کہ رسول لیا ال علیہ لہ یم نے عورقوں سے من کر نےکوتر١‏ رای 
ے سن الودا ود :جلردیم:حر مم 308 
جیا کہ تایا گیا ےک ہت سلرائو ںکا ا بات پراجما دا اتی کت تام سے بن معلو شی کیو ں‌ اب 
بھی ١ے‏ جائ کت ہیں مگ تیب بات ہہ ہ ےگشیتو ںک یکنا بوں می ان یکی کی احادیٹ یش ا سے مت کی طرعت ٠‏ 
متقول ہےگریمیتو ںیا می ہکوہ نشصرف کے علال ہونے اص ر کرت ہیں ا کے فضائلکی یا نکر نت 
ہیں اد بچھرمری تم کی بی س ےک شی رات ب بھی مکی ہی کر یکو دراصمل تعفر عھر نے مرا مکیا سے ۔ عالاککہ ے 
اگل خالط ہے حر تع رکوتراممکرن ےا اکا اخقیارتھاہاں انی بات ض رود ےکرانہوں نے جن ط رع دوسرے اسلا ئا اکا م 
کی یس ڑکیا شدرت کے ساجحد ہلا ہے ای طرح اہول نے ملع ہکی مت کے اعلان می بھی بٹی شمروبر کے سا تھ 
کیشش کی ہے۔ چنانیرانکا آ خرکیاعطان میٹ اکہاگ ریش نے سنا ری نے مت ہکیا ہق بل ال یکوڑ ا کیا مزادو گان 
کے اس افلا نکانتیہ یہو اک ولگ ال وق تکی تن کی قرمت ے ناواتف تے دوجھی واقف ہو مینےلہذ اضر تکررنے لو 
صرف ات اکیاکہسو لکری سی اض علیہ یلم کے ایک مکی کرد اب' اگ رشع پک کرت وج تع نے ۱7 کیا 
ینز ا لک ایک ٹفل ارام سے زیاد ہوک اوراہمی نیس ہوگی- 
قرف سلمہیناکوں مکی ہی ںکیرسو لک رسکی ال علیہ نف ا ون تی ات 
دای برا ے یش کے لا ےت عکرد یز ملم) مرو شریف: جلدوم بعد یٹم 364 
اوطاس أییک وا یکانام ہے جھکریگر مہ کےقریب طائف جاندالے داہتائش داع ے اورجس کےکگر دو قیل 7 
ہوا نکی ایی سآ باویکیں ا کو وادی تی بی کے ہیں جب رشان الب رک ارح یکلہ ہوک یا اوراسلا مکی طاقت ۱ 
ےگ اہر ےعرب کے ال عناض رق کےساتے مو ںکرد بات اوطائ یش بن وانے ہوانز ئن اوزشقیف کےکیلو ںکر 
بی غیت ؟ لی اورانہوں نے ودک عقرسا. یوں کے مات ایک مرج اسلاخم کے مقابی ای اع ۸ امیس ان 
قیوں کے لوگوں کے ادا طاس می ںآ شضر تال لی 2 مکی ارت می دہ تک ہوئی شائزو روش نکہا جا تاے 
اورفرز وہ اوطا اورفزددجوازن نام ےبھی ا کو ادکیا جا تاے اتال نےت یکو نکیا اوداسل فشک رکون 
عطا وف مائی نس غز زوم می قصت ےل نو ںکو بہت زیادہ مال واسباب الگا ٹیس پڈراراوٹ ایوس ہار 
کرہاں وق الس اروگ می تک جہن سلااں ے دیا شر سیفن یمادا 
ال یٹقیعصتہ ہہ ناس میں ضلائوں م انید ٠...‏ 
ال تح اتیل بت رم ۵ك,هءهە۵) ٤ماش‏ کے٠‏ 9 0 










[ فیوشات رضویه (طِمٌ) : 
نے تج ےت 2 
سے پیل کیاحد ی تکیاتش ریش جو میا نکیا ایا ےک کل بر مر با کم ہرکے دن وک ہو واں ٌ 
کک کے دن ےرا کم کےسائی ہبےءلہذااب بات نون +ەلٗ درک ربکا یلپ و كَٔ 28 ی 
۹ہس جک اوطاس کے وت رہوگ ے۔ 
رازحری" تن میاں : وی 
۱ طردمں وگ وںکیںنزکہتہمل مل شیک عم بی بعر 
ال دقت مادرے۔اھمار لگ رتلى”ّنْ ال اورطیا ںگ لکل چناج جبگرنل کے نہ ون ےکیاوجر ےہ نی 
یجان سے پر ان ہد ے2( من ےکہاککیا؟ اہ نی ہو جا ” یں اک جن بیچاان اورشیطاان کے وسوسوں ے؟ یل نحجات 
مل جاۓ) لین سو لکرم لاوش علیہویلم نے ہھ مکوال ےت زع فادیا الہ شمیں کر ےکا ا بات دید ى جا ز 
جم یی مےپنفن لو ککپڑے کے مواوضہپرایک یرت کے لےعورت سے تا( مر لیت جھے سار ے 
یعدابن سودنے بی یت ہیی اَنهَاالَذْبْنَ امَنُوا لا تْکَرمُزا طبلی تَا َعلَ اللُّ مد اماظر:87:) 
(اےایمان دالد اہن پاک چچزد ںکواشتقالٰ نے عطا لکیاے ا نلاترام ھو) _ ۱ 
(ہناری سلم) مووشریف :بل :م یٹلم 970 ) 

بیحد یے تک جات پر دلال تک ل ہے چنا الام ل تل اہازز تیگ بعرعل بابازتضو 
ہی ا وراب لیگ رتا ترام ہے ججی اک ہآ گآ خوالی حدیث بھی معلوم ہوگااور پل بھی دواحاد یگ گی یں جن ے 
مک اجاز تکامضسور ہنا ثابت ۶ چگاے- 

ححضرت این مسحودکا ڈرکودہ بالا آ یت پڑھنا اس با تک طرف اشار ہکرت کرت این مس وی فی ت این 
عیائ سکی رح تک میا ہو نے کال جے نیک جع رت اہن ع یا کے بارے ما میا بت بد پچکاج ےکا نہوں نے 
اس ے رج کر یاتھااوردہیھی تد کےیترام ہونے کےقائل ہو گے تھے جیا ا1 یوای عدیث سےمتلو مہ وگااب 
رجی رت این مسودکی بات ہوکتا ‏ ےکاخ ہوں ن بھی اس کے بعداش سے رو ںکرلیاہواوردوی دہ ک ےترام 
ہو نے کے تال ہو گے ہوں اوررییننکن ےک ریس جواز سنہ کے طسو ہونےکاص را گل موم ہی ضرمواہواورال بجر 
ےہ1 ٤آ‏ خرکک جوازصم ےتا ار ے ہوں۔ 

لسہی ونس تشيعخلبستط2 
کہ) جبکوڈامریکیش یس جاور ہاں لوکوں سےا سکیکوئی شناسائی ضہ دی کسنمناکے ہاں دو اپنے قیام وطعا مکا 

0و ۳۱[۔ے 









فیوضات رضویه (طلرہم) بڑھھا4 
بلرویس کرت وا لکیاکورت سے انا عدت کے لیے کا نکر لیت جچنی مدت ا یم نا :دا چنا ٹچ دوظورت اس کے 
ماما نکیا دک پھا لکرتی اور سک ھا نال ہا ل کیا یتنازل؛ولرالاعلی ازواجھے اوساملکت - 
ایماتھم) رتا ا را وکا ڈو وڈ کشر دسکعلادہ رش متا وترامے۔ 
‌) رمزی) 
آیتکا حائمل مہ ہےکہجولوگ ا پش رمگاہو لات یدہیں اورلونڈ ایل کے علادد دوس ری عورنڈں ےتذو ٹا رسکنتے 
اان پالام ٹیس پلنن ولگ اپ دوں اوادڈوں قاع کر تی جک اع کذرہاٹق 
ور پراپنیجنی وا یکا ا می کرت گنٹوو کاطرف گی ہر ددم طول کہ کر 
ترامکیط رف خجاوزکر نے والے ہیں جن کے یقت طامت ے۔ : 
علام رط ی کے ی کہا ارشاد ےقرف ابن ما کامقصمد جا ہ ےک ہاللدتھالی نے ا لآ یت کے ذ ریہ 
پیزگار ہندو ںک تحرف یا نک ہ ےکدوگودقوں سے اپنی ش رگا و نکی تفاطل تکر ت ہیں الہتہ اپ بی یوں اور اپچی 
لوڈ یں تاجن کی ںکمرڑتے پان کے ذر ماپ جس جذ با تسین پچچاتے ہیں اود یہ الیل اہر ہ ےکہت ہی 
صورت می جوا سکورت پرتسلطعا اک نَا ہد ہضتة ودک ہولی ہے اور ںویلوگ ہو ے 7 اکر دوبیوی + ول7 
اس کے اوراگکےے مرد کے درمیان مرا ٹکا سلسل رود ہوتا اور ری تفقہمتلہ ہ ےکرت ہک غورت کے سا مرا تککاکوئی 
سلسلہقائ یل بوتاجوکنہ ودعور گن چندروزجنی ایل ایک تین رت کے نے ارت پر انا نکواں مرد کے جوا کرت 
ہے۔اس لے دوھلوک یھ یں ہوکتق۔ ا سےمعلوم ہواکہ جو نہ کےطود سی عورت ےئنس وچسکین حاص لکرتا 
۱ جتذودان ول کےزروش نیس نے ج نک تعیف گر ×آ میا ری ے۔ کو سج 
اما تر الد بین راز نے انی رٹ ککھاہ ےک جو سی کورت سے نر جلظرتاک یا 
تی اور جب ددبیویی خغ2چرل عیالہ یزداجب ہوگاکردوکورت ا کے لے علال شہون 
شیتوں کے پارنۓ یی پی تی جا گا ہکان کے نزک مد جا ئا پنانچہ بی مشن بات ہکوہ 
رت این عباس کول رن لکرتے ہو تگو چا کت یں ب باوجودیکہ جوازتعہ کے پارے میں حضرت این 
عبا کااپناقول سے رجھرا کر نخابت ہو چا سے اورضر تک کم انشر جہہ کے کک وعقیر ون کک۷رتے ہیں اورا کے 
خلافی کر بین ج ب کہا لیوات موجود ےک جج تی نے ین اک نضرت ان ما مت گر پائز 
کی ہی ںقذانبون نے فرما اعت الا کیک یش نے وو تہ ۔ نو یکم لی ال علی وملم نے تی رکے ون 
متدراوز اد ھھےکاگوش تکھانے ےن فمادیاھا۔ 




















7 فیوضات رضویه(بام) ' 
پبیشہ بھی ش کیل ےحرمت منعہ کے پارے مل اعاد یٹ 
)١(‏ ضرت ربق بین سر وجنی نی شی ال تزالی عداپنے داد سے روای تک تے می نکہددرسول ال٣‏ ایز ۱ 
لم کے سادا ای الم نےفر پا یں نے یو ےا لک چازت دی ےر : 
تحت او نے اسے قیامتکک کے لج مرا مکرد یا ہے بس جس کے پا ان می ےکوی گورت ہوقذ ا ےآ ا مر درے 
اوران سے جوبقم نے یس دیاےن نے( مسلم:جلددوم:ھد یہر ووی-- 
)۲( حر تمبدالیک بن ڑا بن سب وانئی اپ والدنسے ادردداپ داداے روای گر تے ہی کول ای 
ال علیہ ”آل ہبلم نے پیش لن مک کےسا مم داخلہ کے وقت مکاح مت ہک جات دی پچ ر٘مکہ سے دی دم ھے 
آ پیل الیل یلم نے ہیں اس ےت فدادیا۔( تلم :جلدددم اح یٹ 931) 
ا(٣‏ )حضرت اپی رب بن مرو رش تعن سے رفایت ہ ےکا رکے میک اف رعای دآ ہکرنے اپے سا کوٹ ان 
کےسا لورقوں سے اح ہق ہکی انات دگی راو یک ہیں پش او رم ایک ری یم گے ییاںنککہ: ل 
عام رکی ایک لور تکو پا کی جوان او یگردن دی معلوم وتی تی ہم نے اس ےکا ہکا ام ادس ک سا م ے7 نے 
اپ اتی !در ود بی کی لی اس نے یھ دنا رو عکیاکیوکہ یس اپنے ری سے زیادہ خول در تھا امیر سان کی 
پاد وہ ھا کہم رکی ادر سے زیادہ دش یقھوڑىی دن ینک ا نے سوا مر ری میززے سای سے اپ کرای ددم رےساتھ 
ند دن کک تیر خول و“ ا شی دآل کم نے یسلراو ںکوان کےیٹچوڑے کشم نا ٭ 





جس زجطددم: مد ینٹ مم 9329): . 
(۴) حضرت رب ین سبرہ اپنے واللد سے رفا یت کزتے ہی کہ ک ر۴ اللہ علے وآلہ و کم نے شا جک ےت ٰ 
فراا۔) تی سللم: جلردوم بعد ینز ' وو 3 : و ۱ 


تک زان زی پش لایع ےی تام یا: :رای 
بنا ہی سک وو حتاف کی دتتے ج استے میس آف7 دکی نے 







(۵) ضر ت عو بن نز بی نشی الق تایح 
کہوگوں کے واو ںکوائشد نے اندھاکر ا ہے جاک 
یں پچاراا ور ناخ عم اورنادان ہدمی اھر لام 
.ان سے( اہ نعھباس دش یتو ٹی ع سے ) اہن ز ہی رشئی اق تا لن ےکہاتم اپ ےآ 
عم لکیا یش کے پتھروں ے سکس رکردو ںان شاب نکیا یلد جن ہاج جن سیف ال ٹے جرد کرد و ایک 
پس ڈیچھاءداتھاکہ ایک آ دئی نے ےی ےا ہے جر لٹا یلگا ات و ی5 
سے این ال یرد الا ری تفم یں وا دا صن بی او خی“ ا اگیاگیاایٰ 


نی رسول 1ن“ یش عایدۃ لہ لم کےز مانہ یں مت کیا ا“ در 

























فیوضات رضویه (بلٹث) 
وو جح کت 7 و ك- مرداراورخون اور زم کےگوش تک یر پچھرنذرنے 
کومبوہاکرد یا اورمتعہ ےر کردیے ان شباب ن کہا یھ ری بن مہرہاٹھنی نے گی ہے اکی کے با بت ےکبای نے 7 
٥ال‏ یل لم ےزا نہ س کیچ رسلا لی اہ یہ :آ نلم نے مہ ےت خراد ان غاب نےکہاکہ 
نے رت نار دک یٹک راع نس ا کرت اہ حلیم کرش و ج اما ۱ 
تیم :جلردم :یکل . 9836) 
(٦)حضرت‏ رع ن سر لی یی اتی عناپنے دالۂ سے روای تکرتے ہی ںکرسول اض یا علیدآل یلم ما فا 
اووسریو تی بآ کے دن سے قیامت کےا دن کک ترام ہےآو ریش تن ےکوکی نز دی : نے دائیی 
ندے۔(ج جم :جلدم:سدمعٹر 7وو) 
ہے حطر تی شی ادقدتعالی عن جن ابوطالب سے رذایت جک رس( گل اتکی اوقہ علیہ وآلہدیلم نے غمزو 


عون بت کاب مت ہک ری ےت یا وگ دجوں اش تکھانے ےن ریا( سکم :جلددوم:عد مر 38و تق طلے 
1(" 








(۸) حر ت نی تی اقدتعالی عنہ سے ردایت ہ ےک انبوں نے ابن یا رشی الہ لی عنکنورتوں کے عہ مین نل 


مت ہہوۓ متا تفر اھب رپا وا ےائمن ایال بی اولتا لی عہکیوگ رسول انفری ارعلو لب٥‏ نے اس ےت نزو تہرے 





)11 دانع فزماباادر ال گدیتوں کےکوشت ےبھی۔ تیم :جطددوم:حدمعفر 41وضقطے_‎ ٠ 


. (۹ جن ب نٹ نیل اورائل کے بائیغبدالل اپ داللد سے دای یکر تے ہیں وانوں نے جیا نک ایر تی نے ای 

ھپاس بی اضف ےگ اک رسول اڈٹسلی اون عای: لی زلم نے زوانہ جک میں تاج تد اورگر ھے کےگوشت سے تع فرمیاں * 

وت م: ہز نہر 5ی 1" ۱ 

(۱) جضرت امام ز ہرک ڑشی الذع سے دردایت ہ ےک ایک مرح ہم جن داز شی القرعنہ کے پال جھےمط ہکا 
(تتحین رت کے لے نیا ) رسس قرغ رضدہ اتی اعت جات 
کےموققہ پررسولیسلی ال علیہ دلہویلم نے متدکرن ےکیہمافتف بای ۔ کُناوراؤر:بلردرم:حدیعلم 307) 

(١)ضرے‏ یں یی اللہ نہ سے روایت ےک سو ”لی ال علیہ ول و نے ووون سے وہک نواس ایا 
ہے۔ سن ابوداؤد:جأددوم:حد یٹم 308) 

(۱)حضرتہیی بن الی عطالب فر مات ہج سکرسول اوق٥لی‏ اق اید لہ لم نے تہ کے دو نکورتوں کے اتد سے اور 
ات رتو کےاوشت ےنم خر مایا۔ل سح این ملجہ : جلددوم:حد ینہ 8 مزث21) 

( ۱۴) خبدالھز یز نحم رب ین نضرت ہب رجف ماتے جی ںک ہب مج لو دائ یس نول وگوں 


ہے ا صا 
نے کیا اے امہ ہے رسول یں 















فیوضات زضویہ (ملاٹم) 
اف ایل ہ٥ل‏ مکھرس دوری ہمار نے لے عدگراں ہورہی ہآ پےسلی علیہ الم نےےفر مایا چان گودلن رت لیا کر 
کے فائد٭اٹھا ہم ان گورٹول کے پاس نف انہوں نے پابھی عدمتہمقمرر کے من لا سے اارکرد یا ھا نے سول ایلیا 
“یل ہوم ےا کات کر وکیا 1 پیل وف خایہ لہ زلم نے رمیا کر بای مد ت ”تق راوس اورمی الیک پتاذد بائی گی 
: مہرے پا لگا ایک چاو شی اور ال کے پا پھیلین ا کی چادر میرک پہادر سے مد پی لہتہ ہل ا لک ہہت زیادہجدان ھا ۱ 
ال گورت کہا چادرت پا درکی مرح ہے سو بیس نے ال سے شاد یک ھک بل ا دامتہ اس کے پا تھہرا مع آ اق نیک لی 
ایر زم 07 سے مار ہے تھا ےلوگ اہی نکی دک الات د گا فور ےر 
ال نے قیامتت کیل مد ہترا عفر ماد انل جس کے پا کی نہ وا فورت ہوا لککاراستچموڈدے اود جوقم نے یں دبا 
بس سے پآنودائہں شاو( سن این ماجہ: ہلردوم: عد یٹلم 119) ۱ 
)۱٣(‏ حضرت ای خرف ماتے ہی سک ضرم تعر رن خطابغایفہ بل لوگ ںکوشطبرد ین ہد ئ لم مایا ابا شب رسول نے 
ین مر گی مت کی اات دک راہ ےرا قراردیدیا۔ او کرت جس کےیتحاق معلوم+واک یہت ہکرتا ہے اور بسن ہوا یش 
ا لکو ارز لگا یکر پا چاگاولاے جووائیچیادییکالل کول نے ا تر مک نے کے بعد گے 
علال تایا۔( سن ن ابن ماج : جلددوم :جد نہر 120 
(۱۵مسح اور روڈ شی ال عد اپ والرکا ىہ با نأ لک تے ہیں یں نے جع تج شی اڈ رع نکوحترت این خوای 
شی الف کی بات میا نکرتے ہد سناہے جب نووا و چم ات ۱ 
سے کرد یا.( ملین داری :ہلردرم :عدیٹڈ ہر 8 - 
عم تکب راڈ بن ع با رشٛشی ان نے سا کرام نال 07 
مصنفض نے یہ بات ما ہگ ے ماکرام شیاڈ کان بات پااءنا کیا ضہ وا وناے۔ الہ 
باکترا ا کیا جا مکزا ے :حطر تع بدای نع ا رش ما کے پارے یل ہبددایر ول ہ کرد ہا کو چا ئزقرار 
ہے ےہ ا لکا جواب مصنف نے برد یا ے: ا نک جو[ محضرت مدان ین اس دیی ا ہنا کا و ان 
تففرات کےقو لکی طر ف یی سوا گرا شی ادڈششہم ےق لکی رف رج ںکرنامتنرطور رایت ہے لہا جب ان کا 
بھی جو خابت ہوگیا ان اتد ہز جا ےگا درا کرام شی انڈ ہم کےاجما کے مج مس ا کو ا ق ار 
دیاجاےگاذ ۱ ۱ 
جب گاڑنے میں ای پش ویو دکا طرزوطریقہ 
اصو وفروی با یکا جب ای تق مالک رات سس سوشتو اروا عمال 












فیوضات رضویه (طارم) 


ری کت ہداس یچ ا جات ہے ۔ک ضر رم یبودوقصارگیانے اپ اذیا نکو بل ڈال اوران کےا لام 
دی ےٌ کر ہے نے ای رس اب شع اد ناس اسلام کےاعکا مکانقہ رگا کر( نو ذ بابش )اسلا مرش مر نے کے درپے 
یں کن با مہ بکا اجار اودالا مکی تفاشی تکا ہبوت جوت ہےکہ یرد بن قامت کے ون تک سلمافوں کے پا 
اپ اسکیصورت مر ےگا وا ومسلرا نکیل ہی کیو ش ہو او رقیا مت ال وش تت ہگی جب اس د نیا ےآ خر جکنہ 
شریف پٹ ھن الا ہوگاادرو٤وصال‏ نگ جا ۓگا- ۱ 
نیا موق کے بارے مرفْتی بیان 
پڑوالیٔگاخ المزَقَُّ اط لہ بن ْتَِ رع را دیو کامکٹی یل عَقَروم - 
َال رر رَحمَۂ الله :مر صَیِٔخ لاملا الیکا ع لا یل بالشْرُرط القَايدة وَل 
ا آنی بتمَممَی الْمنْعَةوَلْييرَة فی الكقردللَکدیی ء وق تق َا ِا کالٹ متَۂُ 
التاقیتِ آؤْ قَسْرَث و الناقیت مُو الم اِجَة المنَْوَقذ وُجة ۔ 
تج : ۱ : : 
ےت وور'موقت یا '' اٹل ہے تی ےکر ین کسی عورت کے ساتخہ دوگواہو ںکی موجودکی جس یں دن کے لئے شاد 
7 ے۔ امام زفرفر مات یں :ری درست سے اورلازم ہو کوک نیا پافل الا کی وب سے انی ہرگا ہماری دیل ہی ے: ٴ 
ا رہن نے تدم مفپوماستعا کیا ہے اوزکق دم معن کتبا ہوا ہے۔ائس بارے می کوک فیس ہوگا موی در ت طول 
ہی ے پافقرہوتی ے مرو دق ت کم نکردیناح کے اقیار سے ہوتا ہاور چزبہاں پا جادیاے۔ ٠‏ 
ال پش کےتن رک :کا مق کی ایا فکایالنا ۱ 
ععروف شی رصن مب رھت ہے ۔اگرخودکورتاورمردچا ہیں خی دائی عق دکاصیذقدکیمدت اود ینکر نے کے 
بعد یک ہیں اذ ارت کی "َو تی فی عو لعل اتور لغم اود کے برق 
رر یس رش یں رہ 
مر کیل ے کے "ہو ج|ٹ موَت تی مل فی الت و ناد ھنی الف فلز * بیرف مولات 
سرشق ہے بش ال کے" :قلْتيِمْرَخی گا "ۃعتر ءا( خامتی-ط۳۳) 
اح تاداع مواقت می اد فرقی ی ہے :فا مو قالطا اماک ذر ےق ہوا ےر پیش نظ 
دقع تال ہو ہے چان دونوں کے ورمیان دوسرا نیاوی فرقی بے :فا تر کواہو ںکی موجو گی ش یں ہوتی 


چیا موت م ں گواہو کی موجودگی شرط ہوئی ہے۔امام زفر کے نزک تکاح ضوقت درست ہوتا سے اورلازم سھ جات 




















فیوضات رضویه (یلیٹم) ۱ 
ہے۔امام ذفرنے اپنے مق فک تا ئیدیل بیجن کا سے :ذاسدشر الا کے نیج میس نام لام ہو جا ہے اورش کا لعزم ہو جال 
ہے اس لے بیہا ںچھی ان کی شر کوکا لع قراردیا جا ےگااو زا ہو جاف ےگا اتا فک دیلی ہہ ہے :یت کامفو رکتاے اور 
اصسولى ےکن رٹل می کانقیارکیا اتا ہے۔ یہاں مصف نے براصول با نکیا موقت کاٹ مدت کےک یازیاد: 
نے ےکوگفر کیل پڑت وو صورت م نہ ال ہے ا کی و سی ہے : یتر کرنے مل ح دک فرمت ال بل 
ہے ادددہیہاں مو جود ال لئے ا ےترام تراردیا جا ےگا 

: می مقلدین کے ند یک اجکی زنابرعدم عدکایان 
ارت دیگرزناککرنے پرھذنیل ادود بطامی شش جب لا نہب خی رمقلدی نکافرق بدا ہوا ت انل فرقہ نے شووت پت 
اھر اپ فرقہ می شال لکرنے کے لے یمدق سکوع کے نام سے ز۴ یھی ھی دے دکی چنا ران کب ے پوے 
نف علام دحیدالز ما شش نے ق رآ ن اورححاحع س کات جمہکیا ہے نے صا لود یک ' مدکی ابا ت قرآن پا ک کال . 
آ یت سحثابت ے "(فزلالارارن 2ج) 
جبکقرآن اک ے مت تل رض لاب ناورپ 2 کوسزا'' مات زی کا کیا کر *ءانہوں نے صا فا( 
پل لک کس شی کاراب :لق ای کہ ےیترکیکل می شک تر رک رج بکرعدیانت و ہکان ی کے اننا ابی خر 
رفا ال سے مل ک گمرکےشرفاء چی کہ برض فرقہ ہے جس ن ےگ رگ ھربیکا شرو کرلیا ہے اب بب ہت بر لان ہونے 
اون نے سوچ اک اپنا کم چاری رگھویکن بدا مرتقبو ںکوگروت کرو دجیں رہ کک یس اہو نےشریارا ایب 
می پھیڑاجرت زےکرزہ اکر نے پر کی ۔ال ایک جوالے ی لکقی بےےایماغیا ںکیل۔ 
ایک یش ددخوا جن کے اتد فا کاگم ۱ 
(وَتیْ وزج رای فی عفةووَا تو رَختامت ليَسل لغ َکهَا صَع یکاخ ایی ۰ 
برجل یْكاخُها وَبَطل گا لخغری) لا مل فِيْ ِخْدَاممَا ء پۓتلافِ مَا إِذا عَمَم 

٠‏ تق خر ز یل کل روہ ةوکز ل ارب الفرِمَرط تہ 

“تم جَْ : جَییٔع الْمسَمٰی لا ُ 

عَلی مَھُر ِنلَيْهمَا وَھیَ مَسْالةالاضلِ ۔ 

تیم 
"مود رھ نےۃ مَيسيسف سڈ ۹ئگكکكکٹٹ۶ > لئ جائزثر 
ذ ا کین دک ا ئورت کے ساتھ ا ہوگ ٹس کے ساتھ ا کرای کے لے انتا تاور دوس کاکورت کے سای 


عادهھو 


یگاُها ئة لی عیرس للا َمٰعد ندم 

















فیوضات رضویه (بلم) 





و ام و چس شا وی 


ایک ؟ زاجٹس اورک خلام ‏ سکوا ایٹھیخ ید لیا ہے کیوکگہ فا سدشرائ کی موجودگی مس سودا ال ہو جاجا ہے اوراس سودے مل 
زا روا لیک ناش رط تھا( برکود و یالاصوزت میں )فان شدوقام برا کورتکو ےگا ٹس کے اکا حکرن جا ھا 

بیماممالوتیفہ کے نز دک ہے ۔صا تین کےتدنیک یش ویر مض تاب سان دفو ماش ہے 

گ٤(‏ ضف فر مات ہیں کاب ا٥ل‏ میا )ما سٹرے_ 

عودرق ‏ کونفاج یش کن کی مات کے ذدال ٠‏ 

دددگورٹس جو دوس رکیگورتوں کے سا تع ہوک رح مات می سے انی ہیں اوران کی تھی ہیں _(0) اشٹی حور ںکوش 
کرنا(۲) زوات الا رعام گت خکرنا_ 

یت امت یشنی اشن عو رق ںکوشع کر نے کا مطلبِ یز ےکیش رمع نے جس راو لک ا ات دی ہے ان ے یا رفا 
کرنا چنا یش ریت نے آ زادمروکوایک وقت یں نپا رکا کک اجازت اورغلامزایک وقت شی دولکا کک ا از ت دکی ہے 
مبذی؟ زان کے لئ میا ئونئیل ےکر دو ایک وت من جار سے زیادوودتںکائ عکرے( شی ار سے زیاد گور کات 
یدگ جناتۓ) اورغلام کے لیے می ازس ہےکدد ایک وقت میں دو سے ز ید دکورقر کش کر ےآ زنس کے لئ جائڑے 
رود ایک وقت می پٹی چا ہے ایام باخد یاں کے باندیاں رک کی تنداد یکوئیقی یس کن خلامکواغی راع انی رکا 
رن جائزڑیں ے۔ا ار اکا قااجازت دیدےآ زاس کے لے چا کرد یک وت چاوقں ےنا زسکتا سے اوروہ 
انور خواہآ نزادہوںخواہ با ند یاں ہول او رآ نراددوٹو ںی ؟ یع ہیں۔ 


ایس نے پا عورقوں سے کے بعددیکزے نیا حعکیائ یل چا رکا شیا جائزاودپانچو یکا ہال ہوگا الگ پانچوں “ 


ے ایک حی عق می نما کیا پا چو کا نیا با ہدگاسیط رح اکر خلا نے تن ورتں سے نا کات ینیل وگ یک 
شون نے ینان مرن نکیصورت میں نو بی دوفو ںکا اح ہو جائیگااورجیسر یکا اشل ہوگاا ورگ رون ے 
اک دی عقدمی نیا حکیا ۃ تیوک نیا اش ہوگا۔ 

. اگرڑس یم یکافر نے پان کا فو گورنوں ے ا اود پر دوس با وں یں یٹ رسلمان ہگ ا 2 
نیا کے بعد دکجرے ہوئۓے جھ کی چا یدبا چا تی لگا اولیا نین یدگ سے چنا کرادی جا ےکی اوداگر یا نجوں نا 
ایک ی عقرمس ہو ھت پا نچ ں کا کا شنل جو جا اوران یا چو ےشو ہر جدال اکرادگی جا ۓگیا۔ 

اک ری ورت نے ا ایک عق د ویر دوں سے کا کیا اوران یش ےآ یکین کنا ش پل سے چارفو رت تن 7ۃ 
ا سک اح ایی دوس یخس کے ت بج ڑگ( نس کے نیا یس پیے چا و یا ںی ٹیس اورا/ ران دووں کے نیا یس پچ 
ے پا یدیاںنلیاانش ےکا اک یھی اح مس او ترفیر خی و یا سی کے امھت نہیں ہوگا۔ 




















[ فیوضات رضویه (جلٹم) 
ذدات الا رحاش کر تن گنی لوم 

کن ےکی دو راس یی ذوات الا رامش کرنےکامطلب یہہ ےک رای دوشورق لک بیک دقت اپ لامش رکرا 
جا ۓےگا جآ می ذ می ڑگ ادڈھی رش دارہوں چنا خچردد ہجو ںکوجیک وقت اپ پیا می رکھناترام ہے ای مر دو ببنو ںکر 
پاندگیا :ناکرا نے تاعکر ترام کرد لوہ نکی مکی ت یش ہوں دفو ے جا شکیاچا ال 
یفیل) گے ری ہے نووو ادوو ہق ینیل ہوں یارضات کنل ہوں_ 

اس بارے میں اصول اورضابط رے انی دونورٹش جاک مر نکش فان ار و گر انٹیل ےکی 
ایک کومردطر کر جاۓ17 آ ٹیس می ان دوفو ں کا نیا درست نہ ہوخوادوورشیزھیعقی ہو بارضائی ہوا لی دوگو رت ںکو پیک 
وت اپنے لیا میں دکھنا چا نیس ہوتالہذ اہنس طر دو شقی با رضا گی ہو ںکوشحخ کنا ام ہے ای طرر لی اددائ لک شی یا 
رضاگی پھونچگ یک یک ذقت اپن اش کا٣ام‏ جاک ۷ا۸ ضر خاطس ۷ض رس ۱ 
پیک وت اپ فاںآش زا2 وئیں ہے۔ ال یور ت ت ادرک کے لیے خاوندک یلک یکوجو اس عورت کن سی ہے ) 
بیک دقت اپ نیا یں درکنا جانتڑے اگ را ئود کاڈ کریا ات اس کے تو ہک انس لڑکی سےا کوشا کنا 
جا ہڑگاخلاف ا کس کےک اکر ا ٹک یکومردفت ضکرلا باے تال کے لئے ای ئورت ڑا با پکا ون سے کا کر 
ایل ہؤگا) ا طر عشی اوت اورا کی ین کو ہیک دنت اپ ام 0880982 
۰۱ 
0 


کر کے سےا 


َوَمَنْ ا٤ٌعَث‏ عَلَيْيه امَراة آَنَه تَرَوَجَھَا وََقاَ 





الْقَاضِی امْرَآه وَلَميَكُنْ 
تَرَرَعَيَ وَعَه الْسُقَام تق رَآن تَكَة بُعَيمها 4 رَسهاعِنة ای عٍ 7 وَهُوََوْلَ ابی 
یُوْمُف اولاء فی ںہ لی وَهَُ فو محمد لا يََۂ ا رز التَاِمي 
تاس ياَس العمَةرۂ نھد كبةَتَصَز کا کر لم عِہة از مار 
: وَْبیْ عَييْفَة/] النْھُوۃ للع وَمر الْسْجُِتَعٹرِ لزثرفِ علی عیق: 
الهَدق بشلانی الْكْفْر وَالرقِ رن الْإقوت عَليَهِمَا مُتیْیْرٌء ء وَإِذًا ابُعتی الْقَصَاءُ عَلَی 


َ‫ 2 رس ے 


الْحجَة وََنْکكَنَ تَنَقيده بَاطِتا تق لگا نفد قطَمًا َلْمَارَقَت یخلاف انار 





لْمْرْمَلَونٌ فی السْبابِ ت تر رَاحُمًا فلا امُكان ۔ 


ہے 














فیرضات رضویه (لاثم) 
تر جم 
۱ خرس تفلا فکوکی عورت ہی دنو یکر ےکا لفن نے ام عورت کے سا شمادگی کا سق سور فرےا تی 
یٹ کرد ےاورقاصی ان سور تکوائ کی ہیی قرا قراددیدرے عالانگہا پش نے ئل عورت کے ہیاتدشادگ شہکی ہق ددکورت ال 
مردکےس اتد وی بےاوراے انام رات لح تکر نے د ےک ٤ے۔‏ نگ امام الوفینہ کےفز کی یک ہے اور لے اماماہولیسف 
بھی می را ےی سان کا دد راقو لی ہہ ہے اد یی اما خھکی؛را ۓجھیا ہ ےوہ مردالعورت کے ساتھصحب تن نی کرت ۔ امام 
شاف کی ا بات کے انل ہیں یں سا لک وہ ہے :قاشی نے وت کے سوالے م رم کی ہے کیک یوون نے ا کے 
ات جھوٹ بول تھا تمہ پالکل اسی رم ہو جا ےگا یی ا (قضی با کے ساس مہ بات مہ ہو جائۓ دہگواہ لام تھے یا کافر 
تھے امام ابوعفیفہیفرماتے ہیں :قاضیا کے نز دی کگواہ جے بی شار ہوں گے اوردچزجت بے دگی کیک سپا یی مق پٹ 
ہوا گان بن ہے چیکفر خلا ذی پش ہونے انس سےخلاف ہے ان ددنوں پہش دا1 آسالناے۔جب' ای کی نیاغوت 
پرہواوراسے پاطنی طوربرنافکر کن ہنی کا کو برقراررکن' "الف مکرنے کے لئے ررفیصلہناذدتورہوگا ۔ یی ولاک 
مرسلےکاجم اس کے برخلاف ہے سو تی دس ساد 
قضاءءقاشی کے گا ہرادا طنانغفا زکا مطلب ٠‏ 

نس لوک خی اورجلد بازی یش یمج لیے ہی سک شا *قاضی کے ا ۶ی 080888" کاو 
نیس ہوگا اوران تعاٹیٰ کے بیہاں ان ں کت پرال ے بازپ لگ مگ ۔ج بک یرامامالٰوطی کا موقت قلد ا ینام 
اوعفی ہکا موقف ہہ ےک ای کٹل نے غلط اوھوٹ وی کسی عورت سے اکا کاکیا۔اوداہٹی حا یرٹ دویھو ےگوہ یی 
کرد یئ ۔اورقاضی ن بھی اس عورت کے می کے موجہ ہون کا فی گر دیا و اب تا قائش کی وجہ سے دوگورت ال لک موجہ ُ 
جوا گی اودائ من کی استتاغ ئل ہوجاےگالیکن اس کے سا ساتھھاک پش سکوجوٹا ذل کرنے او رو ےگوہ شی 
ہاگ ۱ 
تضا مقاضی کےا ہرادباطنا نذا نکی شریںس ۱ 
قازقاشی کےا ہرد اتا نا بک یی یھی ہں وی ا ےلاو7 زی پچوڑ ایا ےک جس موا لے می جن 
پاے ٹھگ دلو کرد یاو جو گوائ پیٹ یکردے زاس ےعلق سے تضاء قش کانابراویاظا نفاز ہوگا۔ تضاء قاشمی کے 
نیا ہرادا طنانفاذکی شی ہیں 

لی کاو فص حق اوخ لتاق ہو یکا کو کا عق ہوہلار یکر نے الس سے میا ک یھنن کا وی 
ہو تلاکو عورت ڈو کر ۓےکمیرےشوہرنے جھےطلاقی دے دگیھی ا ہذااک تقد وخ کاؤگوی ضہہوق تضا ءقاشی باطن از 















فیرضات رضویه (جلم) 
نس مگی۔ 
لاک رس نی ۱مم ۱ 
1 (۱) ملاک مرسا کا وگوکی ںہو اک سا مب ہی کے ار ملاک کو کے 

نککیت ج ںآ ن ےکا سب بیان شک ے الی الا ک کا اک م رس کا جات سے اہ اگ رکو خر ض الاک مرسلکا دو یکھرے 
اورقاشی نس ک ےن مس فیسل۔کر دا ضا وقامشی نا ہرا نام ہوگی با نا :ایی گی ۔ ُ 

۱ )۲( 

”حا لمہ ا +کا اعحال رکتا ہو شی ا با تکااشال دک دہ حقد اب قائ مکردیاجاتے ۔ہمشا اع اوراگ رد معالمہ انتا ۔کا 
۱ اتال کت وق سرت میں اش یکافیصلیصر فا ناف ہوگا۔ ان :از ہوا خلا مرا ٹا : وی میراث رفار 
رٹل ہد بال ہییاددال یں دو ہار واشا کشا یہ یں تا ۔مخااکو یٹس ہبوٹ کر ےکہییدکار ن شھاپےإ 
یس لھا ا وی لے ایارگر: : او زدتی ال پمونابییش کرد ےاورقاضی انس بینہ کے ہطا اق مل ک ےق میس فیصاکررے 
قر ال صورت میں اض یکافبص لہ ضرف نا ہرانافز ہوگابا ا نا ننس ہوگا۔ ال لن ےکرمیبراٹ نے ان رانا بنگره نیل ے۔ 

(۴)وددعاا۔ ''صسحل قابل للعقد'ہوفژیاگمراکریل می ہی قوقو کر ےکی صلاحی یش بات ا فصورت مل 
تقاضی کا پیصدہ نہ ملا ہرا ناف ہوگا اد نہ باطنا_ کو کسر ور کے پارے میں ڈلوٹ یکم ےک بیرمہ گی منلوجہ ےتلکن 
عصورت می اکر وو مگ یگوہ پٹ کر رے اورقاشی فی لبھ یکرد ےن بھی کا فیا ھا ہاور باط سی طرحع ی دم مگ 
کیو محل قابل للعقد ع ان ے_ 
تی نے فیصلہ بین ذ ادن کے نکر لاعن المینٔ 2 +۷ 'ھ ہہ !۳ت 3 












موی طور یر بی ائ را کاپان مھ "تپ 
وٹ یگواہی کے راس اص لکرنے۔ ٠‏ 

! ظا اخرا 2 شا معلوم ہو ےشن یقت کر مرا ے۔ا ای وجہ "وی ےگ نفروفگی دڑتم ئل 0 
و بی اور مو 
خر ضتو ”یڈ کبیا بٰ7 یا الکن ا کا وت نیل ہذادوصرف خیال اود دہ مکی دک حور >کی' 
دس امف رو ود ہوتا ہے جوائدنیشو کی ہذیاد ری قا تم سے بات جبنائلن دہ دقو رذ مہ بت ہیں اوراد مغ دض قائ رک نے 


وا لے ےکی راۓ درستہولی ے۔ 


تھوہر آ 


فیوضات رضویه (جاثم) 


اک شال روں تپ بتروستان 22 ےت ین اممریکاسے نی رمعاب ہک ردپاتھانویا نی بازوگی 
شال شود ایی کل سے ہنددستان امم اتاج اود دس تیگ ربن جا ۓےگااویھی د یا رکےاند یھ ۔ 






ٹن بیصرف خیا لکک یہ مال اموریش ہندوستان نے ام کہ ے اختلافکرتے ہوئے ! پیا اھ مات _ 


ری ۔اکی بفدستان نے اناسب سے بڑادفا گی سوداکاہے ۔اس کےتصو لک امریکہہرول ‏ برطاش بفرل سکوشاں تے۔ 


ا م ام رکید راک اوبااای لیم کی نہ نے خادات وا ج ےہ ےرس کے 1 


شی چانز دا کت مس مود کیا 

امام صاحب س بلق ے اڈ شر چاو لدلد مرف لاج 
ہا۔ 

مصلمانو ںکی ود سوسالہد وت می اقترا کے دردبست شف ال رہے ہیں ظا ہیں تن 
تیوقت اون ری ہے۔ ای ودای خلاف تب ویو مت :نال حکومت ہو مفلحکومت ہو ہیں جار می ١ے‏ * 
کت واقعات لت ہی کرو کال پہت یہد گے تےک ہت ود تاد حا سی ےجو ےکا یکر کےا مامل 


کر لیت ت9خ ما کا کایویی ددرام کسی اوداس کےمقائل میں زاردو رای ہے واا ےل ا مس بای طیل۔ 


دورآدییکے مقا بی بہت کم ہوں کے رای ہ ےک ہا ریہ دوک بات ہے۔ ال کا اص یو سے 5 
خی سکیا جا کا 

جا رج کی ای تاد کین کے انی وو پچ اور خیالایصداقت یقت ےا س7۷ 
2 اک کے طادداام ساب کے موقف بی چند اناج بھی ام فور ہیں ۔ 

یس نکی عورت کے خلا ف وج ہون ےکا وو کرد یااورقاشانے ای ککےتن می فیس اکر دیاتآ آپ نل 
عودت اہر ا لیکی نوس ےکن پ1 ا کی کو میں ہے۔ ا لکامطلب یہ ہےکہتقیقت مل نا کی جوااو کرت پ 
واجپ ے١‏ سس یل کے بعدووا لف کواپنے او قذرت ضردے ا ل ےک تق مر 7 0800 0 
رت اکپ کو اپ او قررت دق ہے اوررقن زدحیت اداکرن ےکی اجازت دج نے 
زوجیت ادا نے نین ق7 ش پاش یک ایت عاصل ہے بای ن ےکیشوبر ماک رت 00 یدگ وکا 
عودتش زوجیناداکرن ےکی ایا ینیل دےدرقی ہے۔ اب قاشی شوہ کت جی یص ہن ےکس اور موی 
نے پاس سے ہاگ مائی ہت قای ا لکوچکڑذاکر دوباروشو ہر کے پا نمچ د گا ۔خس ظمرع ووگورت ایک عذاب 
تل ہوجائۓ ادا کے پ ھی یکو صورتنیں ہول۔ 

اکرش جرنے اس سذ بر دق ؤش یکم ادد یہ پیداہوگیان آ پیل ےرود ظاھراثابت النسب ے حقیقتاثابت 



















فیو رضات رضویه (طر' 2 ۲ 
الىسب ےق سے ھک ساودای عالت تل ج بآ وہ 
عورت ا ما کے پا گا اک رای کورت ے سی اورے ڈیا مکرل اتی صورت 5ا ١‏ ا ںکوزا ارد ےگااورا لکاور 
حا زنا می شار دا لیکن باتادہ نا درست ہے اورا دوس ر۔ ےو ےا کرای کے ہجے ہو ےتوہ جچے ظامراثنابت 
الضسب نیس اور باطضاشابت السسب ہیں می موا مہ وراشت وغیروکائھی ہوگا_ اک ہارب 
7 اوردو ڈپاطناوارث ے- ٤‏ 
اظکامم کے ظا رین لکرنے بی اعد وفقبیہ ۱ 
اکا نا ہر لکیا اتا او ہاش نکامعاط اف چردے۔, 
ا کا جو تک کر سا وت و ا ینک نے ہیں 7 ے‫ 
اس مات ردانہکیا مک سی ے بی تل ہحیرن ہک ھمتیوں یت یئ میں نے 1 ایک دی مارکا نے گیا با 1ال اللہ لیکن مس 
۱ دی مس ہے تر سی سے پاپ ے اس واتی کا ڈگ رکیا رسول ار 
تک نے فرمایا اکیاتر نے اہیپننش کےکہ بے نے کے اوج دقرنے ات ےگ یکردیا یش نع شکیایارسول الڈر نے ای 
جن کےخوف ےکلہ بڑحافقاز ول اللہ نپلگنےف ما یاتم نے ا ںکادل چ رک رکرو ںی دیکھا؟ جس ےت مکو پت پل جا اکم 
اس نے دل ےک پڑھاتا یٹنیس ہرسول اللہ ار برح لمات دجراتے ر تنک نےتنا ایکوش ا شی وق 
اسلام ایا متا )( (ئ سلم: اب ے۳ ء قرب کنب خا ہہک رات ) 
ال آاعدو سے ہت سے مسا لکاا اط ہوا ہے ملا خائ لکرعددد کے بارے می کہ ض بگو ہو کی شبارت پپری 
ئےہو :جال کرت نگواہوں نت ھاکری کک ہہ نے زہانکوں سے دھا ا دثابت ضہہوگ گر چان کوک 
تی بی ہےکزن ہوا کن کو یکانصاب پا ارگواہو ںکا ہے لے حدفابت نہوگا رکا مع ال کے پرد 


کمردیاجاے' 8 


اخ ا . 
رہ خیال شی کی میا ہرہوجائے دوقائ اظٹا سس وت 
ان کاخجوت یہ سے ۔ححقرت ابو ہ یور شی ال ع نکیا نکرتے ہی نکرسول الد ٹل نے فر:ا: جیٹس روزے می ںول 
سے پکھا یا ذو واپناروز وپ راک ےکینگ یا سے ارڈتائی نایا اور پلایا ہے ۔(مسلم ماس بابأان اکنل انی ) 
ای روز ودا ۔ نے بیو لکرکھا ٹیلیا اود بعدییش سے یادآیا اک رووتذروز ودارتھا ا کاروز وٹ نچ ایک بی اہر 
ہونے داع ال ایا رموگی۔ - 





ہے اب تیر 








فیوضات رضویه (طمػ) 
حر تیدام عم ادا انف رات ہیں کا این نے یکو مریگتے ہونے رو1 رھ ےت 
میس پیتۃ چلا چا دنن ہی انا ہے یکا نر ہے یی نے انرعر ے میں زکو دی بچمرائس رما ہرہواکردہ اسکا پاپ ہے یا اتا با 
ان ضوروں ماس پراعادوداج پیش ہے ۔(الجھبرة اکر :ا۴ص ۳۱۸؛:رماعیلا ہور) 
شاذئامیاہکافضول :ول سے پ برک ے٤یان‏ چک 
7 علام امن نی یہار ہک ہج ںکیشادوں فرح طرح گ٤‏ ریس برلی جائی ہیں : رلک میں تسم جرقومد 
خاندان کے روارج اودرریٹتے دالا تہ جو رس ہار ےلگ مس ایی ہیں انم لپن کک رکیا جات ہے ۔رسو مکی بناعرف بے ہے 
لی نبا یٹنا اجب ات اتب ہیں لاج بک کی زی مک ماف ش ریت ے نات ہوا وقتکک ا : 
تام نا جائ کی سکہہ کت ا نکرین ارد نازیادثی ے: نر یقردد ج کرد مک پایفدک ای دم ککرکنا ےک کنل 
تام بتلادمون 
سروں اد قب /ة یںکباول/ ےت یگرر مک چو اگوار یس دش ذالٹکی جوان سے اور 
رسوم اداکہ تےکادد پش و یہن وگال دسو مور اورناں اروا ویندہو۔ اب یسوم کے 2 
کر ےکو پیک جن طرع طر کیاکی کرت ؛ اس خیال می شک کیل سنل نانے لو شاد کہ یی ہیک ارد ٹے ہیں 
بہت کی خراناں پیداہوجائی ہیں ۔بن لیگ ترضس کرو وا دی چیہ الہ کر د ےکن مم 
تسشن لات ون کے پا جیج۔ 
اودسودئ تر کیو یتآ کی سد لین( سط رع ام سیر ہناگی تام حد یٹ می دوٹوں پرکعنت آ اڈ (گزوگل). 
٠‏ ورسول( لی اللہ تزاکی علی:یلم) کمن کے تق وتے اورش لع تک نال تکرتے !مگ رر وڈ گوا نی کر تتے ۔پچھر 
گر باپ داداکیکائی ہوئی ھا حداد ےق أ ہے سودئ قرض میں مکغو لکیاور نرہ ےکاٹچھونڑ ایگ رو رکھاتھوڈےدلٰوں می شور 
کامیلاب س بک بہال گیا ا۔م ائدا لام ہیئ۔ کان نے کے یہی ںگیادد بدرد نارے مارےپفذرتٗ ین نکھان ےکا شی 
ر ےک ای لیس پریکیکٹر تی اکا یھی فرفررک 2 
نمصرار فک ویج ےمسلمانو ںکی بش جا دای سودکی نز رہولکیس :برق رف کے تا تاور کتشد 1 میزاپیہ سے رجی جق 
عزت بھی پا انا ہے۔ بی سارک ای بربادی7ہمگھوں دہ نے جیا را بکھی بت یں ہو کی او رسلمان ابق نول 
خرتیوں ے باڑش1 ت یی کیئاب ری ہوا کی خر ای گی دنائ تک دددوں بآ خرتکادپالالدگے۔ 
۳ جب می اکا ققاق دامازاذہ قالیدٴ 
اک ںی رواج ےکی یارش نک وت تع ہوقی یں اوگاق ول ہیں ہیام کرو 7 جی تام 
ود کاگانا رید برا کور تک آ ہو یو کپ بس کے اشعارن یج 



































وھ 2 

ر2 2 

ت 2 

ان 5 

1 

لٍه پٍ 

7 جح 

ڑ2 5 

1 

72 ات 

7 كڑھ‎ ٠ 
٣ك‎ ۸0-٢ د‎ 2! 
خر زی رک‎ 
. و کے‎ 5 
ہے تع‎ 7 
کت ك۵‎ 2۸ 
۳ پک نع‎ 
٭ال لَ لہ‎ 
2 ۹ ٦ 
ا‎ : 

۰ ڈ 

5 








: 


3 








اعم ت پیا 





ل 
ا 








اوراغلا لو یارا 


تا 
3 


2 
3 


2 





2 


ار یڑ ھتایاضن* 


- 
7-7 


3 بر 
فان ےُ٠‏ 


اود 





فیوضات رضویه (ی) 





و رہہ شھادگی شی یی گے ۔لڑرکی ولا پیل خی لکرح کہ یچاصرف ہو أ کی اولاد ےکا م7 ےگا ایف ینوی ہج سیب ٠‏ 
چوک رک یاگریی ھا لی ہا م اہک یی وہاں اب سی کے بی کاب یٹھکا اد پا ایک مکان تماد بھی سو دی لگا بتلیفِ 
لیو ما ں لپالی می لڑائ لی اورا کا سلسلہوراز پا تھی نمی جک قائم ہوئی ٠‏ شی و لان با 
سی شک موقع ہاو رن تی1 7 کے بعر بیدند نمی ہر ئے بے نک خوش یکر وک رہد ےک رتا ااوؤرصردیٹ نے پابرہ 
جا اکسی عاق لک کامہیں۔ ج2 7 ً 
۱ ولیمرسنے ہے یت اتجاع رسول اللہ ضا تالی اہ لم ول رکروخولیٹ ذاقارب اورد وسر ےسسلرانو ںکڑھاا 
کل 5 پایھلسلران پرلاز) ےکہاپنے ہرک وش لت کے موال یکر ےءالقد (زڈل) ورسول صلی اللہ تھائی علیةم) 
کی خلت سے ہچ اتی میسو بن ذد نیا کی پھلائی ہے۔ 2ہ 

















فیوضات رضریه (بنرئم) 





اوس7 ھا ہے4 


باب الاولیاءوا اکا مکش مطاقتکابیالن 

مصنف علیہ ال رص جب رما تکو با نیکكرنے دائے باب سے فار ہوئے ہیں نو اب انہوں نے را ئا نکاع یل سے 
ولا یت لگا کاجائ شرد کیاہے ۔ کوک اع نام خر مات کاخ تی ج سکومصنف نے ا سک اہمیت کے بی نظ مقدرم کر 
کیاے ہلا ت یا شر ط کک رج می ہےنی ج بی نبا ناد کا کا ہدجاے ہیں یرک ا 
مو جکواخترا٘ کان حاصمل ےکر وقاضیکودرخواست دی ہو ئے مکاح کردا نت ہیں۔ 

مھت کےا ام کےاقیراکام ولا تکو میا نکرنے سے وجود قرف معددم ہوتا ہے۔ پیک اکا مل مونا پیش روری ھا 
لبذامسنف نے ان کےا کا مکی مقدمذکرکیاے۔ 
)انیل 

. علامہعطا والد گن ضنقی علیہالرح کھت ہی ںکہددک دو ہے ج کا تقو ذیصرے پرنافذ ہودوسرا سا ہے پان چا ہے۔ و یکا عائل 
پا ہو: شرط ہے پیراورینون ولینئیس ہوکتا ےمان کے وٹیکامسلمان ہو ناکھیش رط ہ ےکیکان رکوسسلران پکوئی ایا یں نکی 
بو ناش یی فا بھی دی ہکا ہے۔لایت کےاسباب ار ہیں :قرابت ہلک اولا ؛اماصت ۔ 

(درفتا ر کاب الاب یردت ) 

ول 7 یتر یفکایان 

داشرا گی پچ دم رد ود ے 
٠‏ کا کا متوٹی وذ سددار ہوتا ہے؛ یں طورکہ ا سورت کے ا کاا ار اسے حائل ہے 

ای وت پہ اد یناضرورکی جےکہولا یت کسی کے وک ہون کات اکنا وو کرام ہے چنائہیاناپا ےک انا 
کےسلسل ریش ولا یت کے اققتاراس کے ان رش ہدارگوحائصل ہو تے ہیں جوعصیہ جتغہیہول اگ کی حصبات تفے ہوں لان شش 
مم دہ ہوگا جو وراخہ . نل مقلدم وگ پاال بارے بی حصبام کی دو تر یب رہ ےکی جوورا۶ شت یں ہوئی ہاگ رعبات تتقیر 
میں کی خرو ما بول یت حاصل ہوگی پچردادیکو( یہی ال کے ہنس ترحب گور ے) پھر پٹ یکو پیک پچھرنو اس یکو پھر 
ےکی ٹیکود ران مس ےوک طہووق برا وو یت واصل ہوگی کی بہ کچھ سو تی نو ما کی ولا وو( وا ومرر 
یاعورت ہوں )ا تا یتر تیب کے مطاب ا نکی او فا وکواوراگران یل س کوک بھی مہ ہوقق برق وئی الا رحاس مگوع ا اص5 بوی۔ 


ور 





[ فیرضات رضویه (ءل) (4)۳ تشریحات حدايه ( 

ذو الارعام مل سب سے پیل پچ پھریال ولی ہو نکی ان کے بعد ماموں ائن کے بد ھالائیں ان کے بعد ای یٹیاں 
اوران کے دای ترحمیپ کے مطا ا ا نکی او واوراگران یش سےکوئ بھی نہ ہوق تق ولا یت موی لوالا تکو حاصل ہوگا موی 
لوالا ت کے عخ باب الفرال یں مان ہو ہیں ) - 

اگمرضوی الموالا بھی ضہ ہو بر بارشاء وت ولی ہوگانش رط دہ مسلران ہوا کے بحد بادشاہ وت کاکوئی ناب شا اض 
بھی و ہوسکتا ہے بشرطیکہباوشا ہکی طرف سے ا کو ےار دی گیا ہوال کے بحدقاضی کے ناو ںکون ولا یت حاصل ہوگا 
پشرکیکہاپنا ناتب :نان ےکی اجازت واقیا ماش یکو حائل ہواگ اض یکو مات حاص ینیل دگی .را کاکوئ بھی ناحب ول 
ننھیں ہو ےگا 

دای تکاطن عاص٥ل‏ ہو نے کے لیے نزادہونا عاقل ابا ہونااورلمان ہو شرط ےہا اکوئی خلا می کاو یں ہوکتا 
کوئی نا ہنکس یکا نیس ہکن کوئی دوا نی ویش بوسکنااور اگ لی انی ہوسکماءاورکوئی کاخ سی مس ران کاو ہو 
سکیا ہے ای طر حکوئی مسلرا نچھ یک یکاخ رکا و کی ہوناالا یک عا مہب ایا جا جی کوک لان کاٹ یڑ یک7 17یا 
مسلمان بادشا ہی بادشا ہکا نا تب ہوتذ اس عصورت می سلما نکافرکادل ہوا ے_ 
آزادعا قلہ بلک اجازت :کا کابیاان 

ظرَیَنْتَقد يد نا الْحْرَةِالَْاقِلَةالَالِقَة بر ضَاما4 َانْلَمْيَْد علق وَلِیٌ بکُرّا كَانَّتُ 

کا صن ای عريَة ِ بمت ہر )١‏ رَحعَهُمً الله فی اھر الرِوَقة .رَعَنْ 

بت 7 رَحمَ ےن ال لاد ال ری وی میں وَقانَ 

مَاِكَ اتی رَحمَهمَا اللَهُلا بََفد الگا وجار ي۰ لیْمَاء اَصْلَاٌ الیگاع یراد 
ِعقَاٍٍوہ وَالََرِی اِلهرّ مُِلبقَاء لا ا تعَکت رےتۂ از بَری لعل 
َارَة اَی ۔ ۱ 
وَوَجْ الْعَوازِ ھا تَصَرَّكَتْ فِی عَاِصٍ عَيْھَا وَهیَ ِن اي ِگوْھا عَاقَلة مُعَيرَة وھد 
پ الََضَرٌث فی المَالِ وَکھا اعَْؾَار واج ء رن يُالبْ لی بونج گی 

تحت تی الوقاعةء می گار الرزَاة لا رق الكُتءوَر الْکُتء رَلکنْ 


برق ارس بن کر ٹہ وََنْاىٔ ہر ہر 





وف , رَحمَهْمَا الله ناک * 
رز فِیْ عَبْر الْكُفءِ رم کم بن واقع لا رکم وبرُوی رُجْزْعتُعَمَيِ مَيٍإِلی قَوْلِهِمَا 








فیوضات رضوی (ملمم) 


رجہ ۱ 
آزادعاتل اور با لڑ یکا کا ا کی رضامندیی کے ات عق ہوجاجا ہے گر چر وی نے اسے تقد شدکروایاہوفواوو 
لی اکر ہو یائیبہ ہیما مابویفہ کن کیک ہے اور ہرالردایت کے مطالق امام الو لوس ف بھی اک بات کے قائل ہیں - 

امامابولوسف سے بیردابی تجھیمنقول ہے: زاجح صرف و یکی موجووگی میں منعق ہوگا۔ اما حجھ کے زسیک وومضعظ ہو 
جا گا( من دٹی کےاجازت دتے پر)موقوف ہوگا۔امام۷ لک اورامام شا نیف باتے ہیں :اج نکی عبارت کے ذر یج نیا 
مرے سے نعبقدیگڑیس ہوا کیک زواح سے مراداس کےتفصول مقاصد ہوتے میں اود بی مواللہالن خوا تن کے سپ ردکرنے کے 
یچچ میں ان متا ص رم قلل لازم٢٣‏ ہے۔اما مھ ییفرماتے ہیں :ددکل وی کے اجازت دہۓے یتم ہو جانا ہے۔(الے ماخ 
کو چا ئزقراردی ےکی دجہسہ ہے :ال عورت نے خال اپےقی ج تر فکیاہے اوردہ اہ لک ا لبھی ہے کیک دو عائل ہے 
اوربگعدار ہے می وجہ ہے اسے اپنے ماگل بھی تصر فک نے کااخقیارحاصل ہے اوراے شوہ رخق بکرنےکابھی اخخنیارحائمل 
ہے۔د لی کے ذر یچ شماد یکر ن ےکا مطالبہال لےہکیاجا ا ےکراسے ٹیش یکیاطرف سوب تہکیاجاے ۔ پچ رم رر ایت 
می ٹج منقولل ہے :اس بارے می سںکفواورخی رکٹو کے درمیا نکوئی فر نیس ہے نا ہم خی رکفو کے بارے می اعت را کر نےکاتق 
و یکو مال ہوگا_ 

امام ا لیف ہاورامامابولیسف سے پروی تچھیمنقول ہے :خیرکفوی ای اکر جاونڑس ہوگا" کون کے حی لیے وات ات 
ہیں جویشبو ریس ہو پاتے (ی جوعدال تک کم لپ ات )۔ بینی ددای تکیاگیا ہے :اما محر نے الن دوٰو جعثرات کےقو لک 
طرف رع اک رلیاتھا- 
انعقا رثکا حکی دلا یت مل فقہا تا تین کے راہب 1 

امام فی علیہ ال رم اپتی سند کے سا جح کیج ہیں ۔حعخرت عائش سے ردایت ہےکہرسول او ی٥ی‏ الشعلی و ل زلم نےفریا 
جوثورت و یکی احازت کے بضی رفا کر ےا سک نا بای ہے باطل ہے :بای ہے :پچ راگ ماوندرنے انل سے دنا اکیا فی 
پزابرداجب ہوجاۓےگاکیونکرمردنے ال کی ش رمگاہ سے فاکد ایا گان کے درمیا نکوئی بھکڑا ہو جاے نو بادشاد وت ا کال 
ہج کاکوئی دل(دارٹ) ذ×۔یحدمٹض‌ے- 

کی بن سید انصارگ ؛ ٗی بن ایب :فیا ری او ری تفاظا حد بیٹ این جر سے ای کیشل رولی کر تے ہیں۔ 
اوت یکی عدیف می اختلاف سے اس انل بش یک مین عبدللہآہوگوانہ ہز ہی ین معادیہءاورلں من ری ؛الواسحاقی سے وو او بردء 
ےد دابوہ ری سے اودو ہت یک سی اش علی وآ ل لم سےا حد یتکور وایمتگر بے ن٭ ۱ 

ابوبردہ سے دوا لو موی سےاوردہ نیکم سی ال علیہ وہ لہ یلم سےا کی امندددای تکم تے ہیں اوراس می ابواسا کا وکر 


ر ۶ جت ےہا 

















فیوضات رضویه (طم) 
تی ںکرتے۔ بر حدیے لال من ابواساتی س ےج الد بردہ کے توانے سے مرف ا مروکی سے وہ و کے یت سے بی 
ریغ ردای تکرتے ہیں۔سفیان کےٹنع سا بھی مغیان سے د+اہداساق ے و وا بردہ سے اور والویسوی سے روا تکگر تے 
لیکن شی سے می رےنز یگ ادا حا کا الو بردہ سےاورا نکی الدسزی کےجوانے سے سی ان2 لہ لم مرو 
حد یٹ کرد می کے اضیرنکا کیل وہ زیاددت ے۔ 

ای لیے کان تام رادیو ںکاجوالداسحاق سے رواب گر تے ہیں اواسحاقی سے حد یت سنا لف اوقات تھا گر چیخیان 
اورشع ران سب سے یادواشبت اوداحفظ ہیں ۔ لب لئ راویو کی ردایت میرے نز دک ال واشیہ ہے ال لی ےکیٹ اورشعبہ 
دوول نے بعد بیث ال الد اسحائی سے ایک یوقت ش لک ہے : 

جن سک ول بی ےکیشودی ن یلان ابودالود سے ردای کر تے ہی ںک ران سے شعبرت ۓکبایل نے مقیا ن نو وبا سحاتی 
سے مہ لے ھت ہو سنا اکرکیاآ پ نے الو برددے بعد ی ٹک ہت انہوں نے فرنیاہاں ٹیل یا بات بردلال تک سےکمان* 
دووں نے ببحدیث ایک ہی وقت ش شک ج بک دوسرے راویں نے محللف اوقات یی پچ راس ال ابداسا کی راو ںکو 
انی ط رم یاد رک وانے ہیں یش بن ٹیب بیشن جن مبریی کے حوانے سے سک ہی ںکرانبوں نبا کی جواحاد یت جج 
سے چو گفی ہیں دو اسر انل دتی پ مرو سگرن ےکی وجہ سے جتوٹی ہی ںکیوکلہ نی ابی ط رع با رھت تھ پچ رتحضرتہ جا کی 
یٹک ہن یکر سی اش علیہ دآلہ لم نےف اد کے بخی کا میس ہوتا ین ہے 

ال دی ثگواین 7ت سلیمان بن موکی سے دوز ہرک سے و+رود سے وہ عائکش سے اورد ہن یک لی اوقرعلی دنہ یلم سے 
روا ٹکرک ہیں تاج ادا ری رہ یز رک سے درد ےار ددعترت ماش ای ےل را رایت 
کرت ہیں جشرا بھی اہن واللد سے دوضرت عاکشراورادہ نج یکر مکی ال علی وآ لم ےا یکی مس روای کر تے ہمیںبفض 
ححد شی نز ہرک کی ہوالع تیشر مر دہ سے مرو حدیٹ مم لکلاممگرتے ہیں- 

این رج کے ہی سک یش نے ز ہرک سے ملاقا تک اورای حد یت ک ےق بات نہیں ےکا اکر نے بیحدیثٹ 
ردان ھن ۔اہذائی یز سے ائل حد یر ےشن نےضحیفقراردیاے سی مین مین کے پارے می کور ےکن وں نے 
کہاکرحد یف کے الف ناصرف اس ال بن ابرا یمان تر سے روا گر تے پیاس 

اوران کا این جرج] سے سا ینیل ہے ان کے نز دک بھی یضحیف ہیں۔ اس باب می می صلی ال علیہ لہ مکی 

حدی ٹ کروی کے فیا نیس مض ما گرا ول ہے جن مع رین خطاب پگی بن ال طالب یدلہ مال ہا رہ 

شال ہیں بس فقہا ءا لین ےبھی اسی طرحع مروکی ےکوی کے بغی فیا ح نیس ہوتا۔سحید ین یتب بن بصررگی اش رم 
رای یع رین بلح زی:ہ ونیم ان مین مس شائل ہیں سفیان ری اوزائی ٠‏ ء الیک :ید اوقہ جع مارک ءش انی ءا ء اور 
اسعاقی کاب قول ے۔(جامح تر نری ءال مٹ۷۰۹) 
























فیوضات رضویه (ثم) 
احجازت وم کے بخی رفا میں مراہب اد بعر 

ححظرت ای اشعربی رشھی الشرعن سے روایت ےک رسول ا نکی اش علی ہآ زلم نےفرمایادل کیا امجازت کے اروا 
نیس ہوک( سض ابوداو: جلاروم:حدیٹر۰۸٥)‏ 

نمی کے نز دیک ا حدیٹکاأعلق نابالضداورخی رع فک سے ےکس نالڑکی اودداوانی کانائ ال کے ولک اجازت ے 
فیس ہوتاجج بک تخت !ما ش انی اورححضرت امام اد نے حد یٹ کے نک ہرک الفاظ پ لکیاہے چنا نجرد سکچے ہی کرای 
وت کت دنا سے جب کرد مقرکرے اود کی عبارت کے تیاغ مرو ووتاکورت خواوعیلہ ہو رکیل ہد و 

خلام دی کے ہی ںک ال حد بی ٹکونابالغاورغی رجا لہ ول ش مان بل رک ےکی اصورت بیس ) جمپورلا و نےکھ یرت 
اودلمامبوعخیذہ نے کال بیو لکیاے- ۱ 

او ریت عائ تی مہ سک ہن یکر مل او علیہ یلم نے فرمایا شس کورت نے انا کا اپ وی جازت فی 
اکا یا ال ےا کا لا ئا ہے اکا اٹ ہے پک کرش ہرنے ا کے ساتدمامع تک ود کت دارہرگل 
کیونکش ہرنے ان ںکیا شر گاہ سے فا دداٹھایاہے ادراگ سی عورت کے و ہا ہم اختلا فک میں جن سکاکوئی وی نہ ہوا ںکاول 
اشادے( اضتمل) ۔ 

اکا نیا باشل ہے بی الفاظآ آپ شی لی یلم نے ین بارارشادف اک گویاد لک اجازت کےافی ٹا ےکر 
متخبرکیا اوران با کی تکیدفربال ہلا کے معالہ یس وٹ یک اجازت دمش یکو ناد دج عاصل ہونا ان ؛ ال طرح یہ 
حد یٹ اورائیمشمو نکی دوسربی عدشی ارشادگرائی(الایم احق ہنفھا من ولیھا) (ائ کا ما غدکیاجاے ج بک ککرال 
تم حاصل درک رلیا جاۓ ) کے مار ونس ہیں اسلئے نکی طرف سےا عد یکا تادیل میک جال ہےکہ یہاں مرادے 
ےک فوثددت و لک اجازت کے بغیرکندے نیا حکر ہے نذا کا کا بل ہے یا یرک جوکس ناک یالونڈگ اوریا مکاتاپاد 
گا اجازت کے بض رن کر ےگ ا کا ماع اض لہ وگا۔ 

ای کےعلاددیہ با تاذ ای شھاع نی چا ےکہبحد یٹ اورالے اعد یشید فرب ہیکرش بی 
کرای می ملک سک خلاف پلوررٹل انی رکیا اگ کان دیڈں مین کے ہونے می موجن نے کل مکیاہے۔ 

حد یٹ کےآ خرکی جم کا مطلب ب ہ کہ جن بی عورت کے دی؟ یں میں اختاف وفزا حکرتے مہیں اورسی فیلہ بتضن 
ٹیل بد ات تذ وس بکپامعدم ہوجاتے ہیں اورائس عصورت ٹیل ولا بی تکاعقح بادشاودق تکوحاصل ہوا ہے ودنب معلوم ھی ےک 
ول کی مو جودگی می بادشاءکوولا جم ت کان حاص لی ہوتا_ 


(141ھ 








فیوضات رضویه (لرتُم) ج4 

دوہ اغ کے کا شش رضامند یکا شر 

حرت ابو ہریرہ کت ہی ںکررسو لک رم اوشرعلیہ مل نے ف مایا مم( حیدہبالقہ ‏ کا نا شرکیاجاۓ جن بک کال 
کی اجازت حاص٥ل‏ نکر جائۓے اس طر نکنوارکیعورت (لش کنوارى پالغ ) کا لگا نیا جاۓ جبک فلا لک ایات 
حافصل تک پا جائۓ میک نک اہر نے عو کیا اک یارسول ادا کنواری ور تک اجاز تکیسے حاصل ہوگی ( کیو نوا ری ثورت 
تشد حاکرنی ے) آ پیم الع پیل نےف مایا رن کرد ہشوگ ر کو یکنواریکورت اپتة نا ںکاجات 
ماگ جانے پراکر بسہب شر دجیاز ان سے پا تِکرے بل خا مو ر ہت ا کی مر امش بھی ان کا اجاز ت گیا جا ےگ 
(بزریوم) ٠‏ 

ا ایم اور تکو کچ میں جن سکا ما ودنہ ہوخواودویاکر وہ9( پیلبھی ا سک شادی د+ول ھ) خواوشیب ہوک لے ا لگا 

شادی ہوگی ہوادرپ ریا تا کا غاوخدم رگا یا نے طلاقی دےدی+) لکن یہاں ام سے مرادشیب بالض ےد وگورت 
جھ بالغہہواور ا کا پپہلاشو ہر بات ھرکیا ہد یا ال نے طلاق دے دی ہو۔ ٠‏ 

عورت سےا کے اع کی احازت اص لکرنے کے سال یس عدبیث نے اک وکنوارکی اوریب بی ہکا ڈرال فرقی کے 
سا کیا ےک شیب کے پارے میں ریف ایگ یاکہ جن بکک ائ لکاعکم عاصل شک رلیاجائے اود اکر و کے بارے میس با لفاظ یں 
کجبٹ گنال کی احجازت عاصمل د کرک جائےلب اعم ادراجاز کا یفرق ال لئ طارکاگیا ےکمیب "ا بدوگورت 
اپے شا کیےسلسل نیا دوش دحاو سکرئی پکیدوخو دک لےالفاطٹش اپ میا امک رتی ہے یا سےکص رآ اشارات کے 
ذربیراٹی ٹا مض یکا ازخوداگہارگرد تی ہے اورال بارے ش کول خائص تھی کنئیس ہوکی اس کے برخلاف پاکر وش یکنواریعورت 
ہت زیاددشم دحیاکرلی ہے اس لے ون کالفا میں اپے میا اع مکرتی سے اور خی رح اشارات کے ذربی ہگ اٹ 
خائئ کا ظھہارکرکی ہے پال جب ا کے نا کا جازت ال سے پا جا ےتذوواپتی رضامن دک داجازتد یق سے بگزیا د77 
پیہونا ے ٹلب اچازت کے وقت ووز ان ےا ات ڈ نا بھی شرم کے خلا فجھتی ہے اوراپلی خاموٹی دسکوت کے ذرلی ری 
اپ رضا مندیکااظھارکرد اے۔ 

اس حریٹ ےت معلوم ہوا ےک یرت کےگم ا ازت کے فراع انیس ہوتان تا کے یہاں ال بادے 
می پیل ہے اوردو ےک اس مگورقو نک یں ہیں اول عیب بالشنی دویدگورت بل ملک ثورت کے بارے تفقظور 
پتا مل کاقول ىہ ےکر کا یا ا سکیا جات ےشکر جا ننس ہے ہش کرد ما جلیہوجنی د یئ مواگرما ہن مھ 
و کی اجازت سے ا کا نا ہوجاۓگا- 

وم کر پروی وا لی جن ہل ہراس کے پارے می یھی تا لا کا تلود یٹول کرای ک ےئار کے 
لے ا لک اجاز تی طروبتڈل بل ص۷مل یک ہز تعافصافکلکے۔ ---- 
ہے .۰ ا 

















فیرضات رضویه (طاشم) 4٥۸(‏ تشریحات مدايه 


خیب صغر وش ود با ہوا کے پارے می ٹلا کاق فو ےکا کاکا ا کا ازت کے اف ہکا 
یکن انی علا کیچ ہیک را کا ا ا سک ا از ت کے اف جائنْ ٤‏ ے۔ .َ‫ 
کر ادگ اجازت نا فق اق دن یکایان 

اما اکرہ پالغ شی و وکنواریی جھہالفہ ہداس کے پارے می فی علاءف کی می ںکہا کا شا ا کا اجازت کے دفر 
انی لین شاف علاء کےنزدیک جائڑے۔ ۱ 

گو تخل سے یہ بات دانع ہوئ یکیتی علاء کے نز دک ولایت کا یدارمخ پر ہے شیا ان کے نذد یک ول کوگور کی 
اپات کے فی رفا حکردہی ےکاضن امیضصورت یس حاصل ہوا جب پک ووکسن شی ببالغ ہوفواوود اکر ہکنواری وو باب یووبر 
ج بک ای خلاء کے نزد یک ولایتکاندار پکارت پر ہے شی ان کے ناد یک دو یکوثور تک اازت کے خی رکا کرد تی ےکی 
انل صورت میں عائل ہوگاج بک دو اکر ہوخوادبا لغ ہو یا نبا ہو لیذ اعد ین خی کے نز دیک بالفہ گول ہے خواوو خیب 
ہو با اکر ہواور تحضر تی ال علہ یمک ارشاوگرائی حدیٹ ولا ٹکیج البکر حعی عستان) (کنوار ور تکا ئا 
کیا جاۓ جبک ککراا لکااازت حائعل دک رپ جا ) شوان کےقول سےخلاف ایک دا رٹل ے-_ 
پپفدکی شمادئ یکر نے کےاسباب لقصانات 

دک :فی کت ہی رقوم سے رود داش رحفرات مل سب بک ناش کر :آ رای ایس کے با تی جن ٠‏ 
سے ا کیم یکر بی اودلکیوں کے اب بافیانقمانھانے پرکیاشتی اکا ممترتب ہدتے یں اسے وا گر بی ات لکا 
ج علا کیا جا سیاصورت :گر ”'لیھلك من عن بینة و یحی من حی عن بینة ' کر لاک پودیل پر ہلاگ ہواور 
جوزددرہے دوھی دیل پر( ۰-کیا ن/) زھورے۔ 
مکی شا دی نیس برای کاصلی حب: 

میری لئ منومات مس اس برائی اص سب دی نکی او رسک مگھرانوں می دی ا عو لکافقدان ہے ہآ ہوارے ہے 
یس جا ن ےرا مکاسلمان ہونے کن کیا ؟ رسلا نکیوں ہیں ۹+ م۴ اورکاف رٹ کید اون ذرق ہے اش 
ملوٹ یس ےک ایک مسکران بش رط ا سلامالل رای ہوتا ہے اورکافر ہوال تکفراللکا ءال کےدمو نکااورمسلرانو کان ے۔ 
اکا رین تلوالكم امام (النساء 101:) * مقین مان اکافرتہار ےکنےزشن ہیں ٭. رن اھ لن 
تو الا صَڈوا عمڈڑی رَعَدرَحُمْأريباء تُْفُوۃَإِلَه بالمَوقة رک رر ما جاء كُم بن العَ) 
زالممتحة1ن " اےاان والر اصر۔ ےاوراپے نو ںکودوست ۔ بناو ہم قذا نکی طرف دوقی سے پا مکی وروی 
تن( قخرآن داعلام) کے س ات جوتمادرے پا 1آ کا ےکفرکرتے ہیں" 















فیوضات رضویة (جلشم) م۹٥4‏ تشریحات هدايه 
برک ےکن ہ ےکر ال کا وک اتا ی کے نکوانادوست بنائۓ او رای کت ر7 آان درسول برا یمان لا نے دی عورت اپ - 
مض میتی الد کےرشن اورخوداہے کن کےساتھزنکیگزارن ےکا عہدد با نکر ے؟' کیااس ےکی بد ےکرکوئی ٹنی نکی سے 
کوک ہیں ایک الات رر آغام رآ رای کے ڈو لک بک اور نے دا ام تک ری ڈال 
دے :زاللة 2 لین اَموابْْرِمُهمِْنَ لمات تِ إِلّی اور َالَِّينَ كقرواأَزلَِا وه اللَاغُوث بعْرِجوتهْم 
بن الُور رِإِلی الیم (البقر2577:) * ال ارک وتھا کی مومنو ںکووٹی وکارساز ہے دواکیں اندمیروں سے رک 
رن ای لے جا تا ہے اورکافروں کے اولیاء شیطان ہیں دوآئیل رشن سے( اسلام سے ) ثا لک اندیرد کی طرف نے 
جاتے ہیں۔ 
حفرت ا میم شی اناجب بیدہ ہوئیں ق مد ری۔مورہ کے ایک رس زار ال شاد یکا پا مت ہیں ءاس وقت ام 
لیم لان ہوپچیں اورا ول ایی تک ہلا نڈنیس ہوتے تھ ببذاام میم نے بیددٹوک جواب دےکگران کے پا مور دکردیا 
کہراے ااطلجہ االلہکیائمآ پک دوحثیت ےکآ پکا با رد نکیا جاۓ ننںشکل می ہیک ہآ پکاف ہیں اور مسلران 
عورت ہوں :او سی مرا نعورت کے لے مزاس بی ہ ےک یکافر کے ساتدشاد کے( مسنداھ طف ضائی ) 
عاا کہا تک سلم دکافرکی شادی کے بدا نکام :ازس ہواھا ری ایک سلمان گور تک غیت اور مز نأ 
دی ےکرا نک یکا فک قوامیت اورگرالی بش دزیاگوا رن لکیا - 


رض کی اد یوں کے موا تفہ مکر نے میں اکی بج ح: 


مر ےتور ۓ کے مطا بقل کیو ںکی اس سی دا درو یکا نیقی بجرمالن کے اپ ہیں اورا نکی ماو ںکوشی اس جرم یش ۔حصہ. 
ملا ہ ےکیوکگہ پاپ ماں نے نل اپ ےگ کاب حول دبیرکھاء تی او وکود تی اق اھ بااور نون وکا ف اتی فی پل با ءا نکی 
سار ےراس اھر پرمرکوز دی ری بل الیم حا لکر نے۰ اٹچیٹوکر یل جائےشن ا طرفتطدا آتجند لان 
حالات میس میرئی بٹیسسلما نچھی دہ جاۓے ےگ یکنئیس؟ ای ررقم دشام دال کید یکرمیری ٹن ڈاکٹ بن جائے :ایر بن 
چائے لکن مین ومسلرا نپھی بے ال کے پارے میں شید یھی سوچابھی ش بوءا نکی پیش رود رد یک میرک یھی ارات 
ا اس کر ےاے اپچھا ٹیوٹ ےلین اس بارے می بھ بھی نو چا اک ہمیرک من یکا اتا دین داخلا یکا بھی ماتک ‏ ےکنیس ور 
عفان می ںکرنہرسے پاس ہو ہگ تخت بر یکا اظہارکیاہوکامارن ےکی دی ہگن نے اھکونا یک ہو 
اکٹ ماتھوں پیل نآ ے ہیں کے ءا نک قاج ال پل مو ز رق پمیر ی گی انکر یز ہان بد لنےاورککنے گ ےکن می 
کی نسوپا ہکا ےق رآ ن جم رکا صرف ت جیا بڑ اد یا جاۓ ول کان تھا یکیطرفدے٭ ہگ تی ذمدارہیںک 
داجھو ےر ہے :ایس یھی پاپ ر ادا کے سولینے جار ےاو ہا انہر اے۔ 

زا ھا الَِينَ آمْرا قُوا انفْسَکُمْ َأهْلكُمَْ تَارا رَفكُقا الس وَالمعَارَق (الْتٌحریم6 " اھان‌وال اق 
















فیوضات رضویه (طٹم) 
اپنےگواورانےگھردالو ںکوا ںآ گ سے پاٹ سکاا ین انسان اورچھرہیں ٠ل ٠‏ 
یک ر پیل کا ارشاد ےج یبن وا تھا ی رعایا ای ذمداری د تا ہے اورا کیا موت ا عالت بل ہولی ےک 
دہ اپئی رعاا کے ساتھ و کرک ر نے والا تو ا تنا ئی اس پر جضتترامگردیاے( ہفاری و کت 
۱ جرذ ا یش ما باپ سےسوالی ہےکردنیایش اس سے ڑا وھک او رکیا یکاہ ےکہ با پآ کی ادلا دکددنیا کی عایشی زنرگی 
مکاح نے وانےامور ےآ ش ناکرا اور خر تک ابد ذزندگی می ام1 نے وا لے امو دی رف کو قوج نہد ہلل رکی حم اس 
سے بڑا وم وگ راد ات دنیاٹ اوس ہے :لہا جھیاپ اتی اولا ودب نکی بخیاد او ےآ شنانئی سکراتاءد یں 
تا تباب دبردہ کےا امنیس لا تا خی مردوں کے اتد اختلا ط وخلوت یس روکاعراشیت سے دو کی رکا یم دوخ وت 
ودای اولاد کے ساتحوسب سے بڑادتوکہ بازاورخائن ہے بل اکر یکوئی خلدقدم ھی اذ دای رسوائی وذلت او خرت 
بی درو ناک ءعزا بکا تنسب سےذیادہ ا لکاباپ ے۔ 
() اس موقحہ بر ایک اہم معاممہ یی قائ ل گور ےکزشرئ نظ رسےلڑک یکا شادی کے لئ اس کے و یک اجاز تضروری 
ہے بگہ جرد ئا جوو کی اما ت کے لشی ہد ان وی شرتی قراد پا نا ہے ءارشا دوک ہے : جوشود تکھی اپنے و یک اجازت 
کے ہیر نایا حکرئی ار ا لکا لا باشلی ہے ءا کا نا اٹل ہے ءا کا نا ال ہے( سن اداد ہن التخری) ۔ 
اک دوسرکی حدیٹ م ارشا دی ہے : کوئی عو تیور تک شادکی شہکرے اودنہ یکول گور ت خوداتی شاو یکرے 
اوروو زامیاورفاشیگور یں 2( یک٤‏ جازت کےار) انا فا خودکرلیق ے( سفن اہین ماے ) 
زایا رای ط رذ نشی ند ہنا چا ٹےکیکادٹ غیزناودلویر کر نے والی کیا ںاگرا کات ارک نی کرت تم 
شرز نا کار کی شکار ہیں اورا نکی اولا ترامماولا دا ہوگی .ا صورت بی ہ ےک لڑکے سے دوک یکورٹ مر کررق 
ہےدوسلان ےجا ن اک رکویلڑک کسی خی لم سے شاد کرک ہے ہخوا و یکیااجازت بیس ےکیوں ن ہو یما ناک ے 
خطر ناک تہ ہ ےکیونک شریی طود پیا اع ال اورم زی کہا یگ لکفراددد ین سے ارق اد ہے ۔ارشاد ای تھی ے ؛( ولا 
ٹوا الشضر بین ختی موم (البقر22717:) 'اورشرک مردوں کنا ای گودق لکوت روج بک ک وہ 
اان :لا لی نیزف ایا :لا جِل وم کا ہم عطق لڈم (الع تح:ة40:) ' یموع وت ان کےنیکازوں ' 
کے لئے حایس اور وکافرمردان کے شی ران و رتوں کے لئے علا کی *۔ لن دفو ںآ تول سے چند چان ہ ےکک 
ممان مور تکا شیا حکسیکافرمردے اس وقتت نیس ہوسکناج بک کفکہدہبرضاو رت مسلمان نہ ہوجائے ولب ااے چاگز 
مجھنا ءاش پر رای بہوناء اس پرموافق تکا انہارکرنا علاء کے مز دیک تفقطور یرکف رادردین سے پیر جانا ہے ؛لہطامحالمہ بڑای 
“ صط ناک ہےہ دولڑکی جوسی خی سلم سے شاو یکر چا ہتی ہے اکر دی ہے اورال کے والد بن اہ لھا وک رھا اس پرموافقت 
ظا کرد ہے ہیں ءآئیس بیدعیان رکنا اہ ےکرا نک کی اور دخوددین اسلام ےل لکر دی نکفرہش دائل ہور ہے ہیں مانتھال 


ون کک ا مہ ۰۰سش00) 








[ فیوضات رضویه (جلم) 


ا ےوعد گ یروپ سے جداموکرانتالی کے نوں اورشیطان کے یوں می شائل ہور ہے ہیں ہاور پا غرجتیوں کےگروہ 
ناوک ہوکرچیھوں کگردوٹش دائل ہوا سے ہیں نٹ اک رما زی ڑھتا سے روز وی رکتا لکن چو اشتعال 
کےےتراممکردوکامموعلا یبد الہ اکا خر سے اوراس کےکف ریا مان لٹ مکااقاقی ہے :زقِك بانهع ْوا تا اط 
اللۂ رَكُرِمُوا ِض تن ماب أکایغ (مر28:) "یا نےکر دای داب اس ےاوں ےافقالگ 

ِ اض کردیاما ورڈ تھا یک رضا مدکی کا نریڈ تی نےحی ان سام مال اکارتکردے۔ ‏ 7 

تک نیشن لوگوں ن ےکفرکیاان کے لے دوز کی اگ ہپس مل زا نک تھا1 ےگ یک د+ھ رای اوردددڈب کا 
عزاب گا الن سے پلگاکیا جا ۓگا ہم پروی ی مزادے میں اورکافر لگ ا( جم ) مم ہیں مریی گےکراے 
جارے پردددگا رج کال نےءاب ہم ایچھےکاممکرمیں کہ برخلاف ا نکاموں کے چوکیا اکر چےہ( لن جواب میں اشنا 
فا ےگا) کیا ہم نم موا تی ریس دی یی رر یھنا رتا ہاو ارے پا ڈرانے دای ناھا بدام رو چھور 
یناو ںکاکوئی ایی -( نا )٣۰۰٢۷‏ ۱ 

الہ اکر کے ات شی علخ اجیارکاالنا ٠‏ 

جریزز پان روز لک رقوعلی لیگ حپرا) اط وی سنا ال 


سر ےگ 


آۂ غیت لور رَةا ھا اڈ یر النگاح لقدم لَخرِنَة ولهةً َكَِس الب 








صَتالَهَ بر انرقا: 

رت حيَا نکمم 0ڈبکزن کر علھ رلاڈ لج علی الشَِرَولِْسْزْرِ 

زی رذ کر از غ تل تک کاب فَسَار کلام رك مرف فی َال . 

رک یك الب قبس الشتاق بِرِسَافا الا ملیف مع تل _ ۱ 
تھی ۱ 85 
کے لئے بات چاو ہ ےک ود اکر ال دا دکرے۔ا بر ےم ام شاک راف بات 
کر :بل ا کرنا اہر ںک ہی ولا سلات ےاوقف ول کی ےکر پوس ہوتا ای لیے 
کا پا کام را سک اچازت کےہشی تی یش لےکناہے۔ .7 

مار دلیل یہ ہآ زار ہے یدوم جی سکواس کے اقب ذق کے کاحی حاصل ٹیس ہوگا۔نابالضہ تر فکا 
جن سکیل می ںک کی وع سے ہوتاسے اوددہڑ بی اوخ سے مکل (ی ٹوو جائی سا ک یىی ناب 
یرف علیہ ے زی شی شاک بی ال اق :نا یراکادا ماف 











فیرضات رضویه (ػم) 
کمرنے ک ےم مکی طر ہوگی۔ باپ ا لکی رضامندی کے سات ا لکام رق میں لےسکتا ہے می وج ہے :اکر ودای ےش عکر 
د ےت اپ ال2م ا کاما ہیں بوگا۔ 

نا بالقغی رعا نہ کے کا میں نرا+ب ظاظ 

حخرت امو یکر می او علیہدسلم یف لکرتے ہی ںک؟ مل ال علیہ لم نےفراا یک اجازت کےبفرماخ 

نی ہوجا(مسندات :ا ئئع تر کی ءابواب الا ج) 
خی کےنزد یک اس حد یٹ اتکی نبال اورغی ماج سے ہے نش یکس نکی اورد ای کا پیائ ا کو کی اجازت ے 
یں ہی ج بک رت امام شاف اورنضرت امام اتد نے عدبیٹ کے نا ہرک الفاظ بن لکیاہے نجرد کے ہی کنا ای 
وفقت کا ہتاہے جب کرو خقرکرےاو رت کی عبارت کے تھا نزیس ہوا گور ت خواوامیلہ ہویاوگیل ہو- 
علامۃبیٹ کے ہی ںکراس حدی تکونا بالۃرادرغی رع قلہ نول نہ ما ہم رک ےکی صورت میں ) ٹلا ر نے اتپ 
اودامامابوعغیف ےأقال پگو لکیا اج 

)١(‏ این عیاس شی ال عنفرماتے ہی ںکرحضرت رسو لکر یی مکی ان علیہ دا نویل نے ارشادف مایا ج غائ نکنارین ہو 
دن کا اس پر(ز رت قکرنے کا) میا مکاکوئی یس ہے اورکنواری لی سےاجبازت حامل کے کے الک ا ںة/اچاہے 
۱ زا سکی خا موی ا س کا اق ار ہے۔( سیضائی:جلددیم:عد یٹم 11768) : 

(۴) رت ابن حا دن اطع فریاتے می ںک رت رسو لکری مکی لی 71 لہ لم نے ارشھافر با ا دہ خا نون اپ 
شی اپنے دکی کے انار سے زیادہ زار ہے۔ او رکنواری لڑکی سے احازت حاص٥‏ لک کے ا کا ہکا کیا جائۓے یا کی 
خاموٹی ا کی اجازت پردلاللتکرنی ہے۔( مض ضرائی: جلدددم :حد یٹلم 1174) ٠‏ 

(۳) حضرت الد ہریرہ ریت العن سے روایت ےک حضرت رسو لکر می مکی الشرعلی ہد یلم نے ارشاوفر اٹیب( شی جس 
کا پیل فکاح ہوکرشو ہر سے خلوت ہوئی ہو ) ام کی منظوری اوراعبازت کے بش لکرن چا ہے اورنہ تی یکنواری لڑکی سے 
ات کے بفی رفا کیا جاے۔حعفرات سا برکرام نے عون کیاکہیارسول الڈ٥ی‏ الف علیہ دلہ ول مکنواریلڑکی ےکس طر یقہ 
سےا جات حاصل لک رن چا ے1۹ پسلیالرعلی ول ےلم نے ف مایا لک اجافیت اومتفودی ا لک امش رہن ہے۔ 

زس ضمائی:جلررم:عدمغنر 1179) 

()حفرتہ وا تد یقہ شی ارم نہا سے روا یہت ہ ےک ایک دن ایک جو ان لی میرے پا کآپ او ریگ لکھھرے 
دالمدنے میرا لاح اپنے بھائی کڈ کے سے ا وجہ ‏ ےکردیا ےک می ری ور شی ہھ سے شاد یکن ےکی بے ) ںی 
رزام ٹنم ہو جا ےکی اوردوکھی لوگو ںک نظ یش ایک باعز ہٹس بن جا جم بکمرٹ ال لکونا پک تی ہویں۔ یش نے ای 
چنا اق یہ جا اور رسو لک رم ٥ل‏ علیہ دی ول مک تا رکرد۔ چنا خیحفرت رسو لکری می ال علی ہآ کت ریف لے 
. چت تھے 














ہر نے حخرت سو لک رم ال علیہ لہ یلم کے ساےن کیا۔آ لی الفعلیہ :لہ یلم نے ا کے دال روطب نرمایااور 
سکی لک یکو خقیارعطافرماد ال پرلڑکی نے عون کیایارسول اوشصکی اف علیہ لہ وم میرے دالدصاحب نے جو پچموکیادہ بھ وک 
فور بن یں ال سے داقف ہرنا اق ہو ںکیاخوات ای اس متللہم رات مکاکو لن ہے با ؟ 
(سننالی: جلددم:حدیٹ مر 1182) 
(۵)حفرت الو ہریرہ زشی ابر عنہ سے ردایت ےک ہرسو لک ری مکی الش علیہ لہ یلم نے ار شاف با یاکنوای نکی سے ال 
ینس کے بارے میں اجازت اوررضا مندگی حاص لکرنا بے اگروہ خاموش رت2 ال لک اازت ہے اورلگرایارکردےت 
اس پس یت یز یر دیس ہے۔( سن ضائی:جلددم :عد یٹم 1189) 
ری شادی ےتا نت یف ریہاوراخلا یگ 
حضرت الو ہریرودے ردایت ہ ےکرسول انڈ صلی اللرعلی ول یلم نے فر مایا لی ےکی فیا کے لی ا کی ا جات 
لی جائے گر دہ امش رتو یا لک رضامندکی ہے اوداگ رووا اکر دےقر اس پکوئی بیس اس باب شی الو می راہ نگھر 
بھی رایت ہے ام خر فرباتے ہیں عدیٹ الو ری جسن ہض ال نک رفرماتے ہی ںک ا اکر یلک یکاہ کی اىیازت کے 
ڈیا حکرد بات یوتف ہے یہاںتککہدہبا لغ ہو جا پھر ام سکواخقیار ہ ےجا تو لکرےاوراگر چا ہی ض حمکردے 
ضس جا لین وخی رہ کابھی می قول ےپ علا رف بات ہی کرٹیم لک یکا باوخت سے پچ فیا کر ایس اور ہنی کا یں 
اقیارد یا جاتڑے۔ہ فیا ٹری شاف ءا وردوسرے خلا ءکائی تقو ہےاما ماحدہاوداسحا کت ہیں لاگ ریم یکاخ سا لک مر 
یا سکی رض مندکی ے یا عکیا گیا جولی کے بعد لکووئی ار اتیل رہتا۔ا نکی مل حعضرت عاکشرکی عدیث ےک 
یکر صلی ایل علیہ دنہ لم نے ان کے ساتفوسا لک عم رح خب زفا یذ ادی ہمعفریت عائفرمالی ہی ںکہاگرلڑ کی مر 
سال ہو ول جوان ہے ۔ل(جائم تر نٰی: جلداول:حد یشنم 0109) 
احناف کے زد یک عاف بین کے اخقیارکا مان 
شرلیعت نے یا ںکوعاق رین کے افققیار تلق رکھا ے۔بردوور کی رضامندی سے می اح ضمظ ہت پل رشا 
اورعدم رض اقلب کنل ے ,جس ےآ گاوہونادوسروں کے لینک نیس ۔ای لیے زان سے انار امن یکویا کک 
معقرہنے کے کاٹ یھ اگیاے اب سوال مہ ےک گنی مردیاعورت سے بر رض من دکیکاا ظا رکر الا ات کیا لام 
مضعقرہوجاۓگا؟ _۔اس لے می نیک تطظر ےک اک راو کے سات ھا رگ رقبو لیت کے الف اکہلاد بے چا میں بھی نا منعتدر 
جا تاےےاوراس سے ماکاک دلو ںکاایک ع عم ے .رظ رہ کےعداد و دوس تہ رای ہے۔ پچھ رن 
ہام کےنزدیک دم یکو اکر ولک یر ولا ای حامل ہو ہے مان کے یہد ےگا کی رضامندی کے بخیرول یکاکیا 


























فیوضات رضویه (ملثم) 





ہوا نام ال کےاوپلازم جاءاے- 
اورفیص کیا اگ اس رک پا نی اقبارسےمنعظ ہت جاجا ہین اولیا ایک لکا اکا بکرن لھا جا میں _ 
اگ را سر کا حکرودں ایال اس پرداشی نہ رد شیا کا مطال یرک رق ہے اورقاشیش ربیعت ا لکا نا مرج 
۱ ا ںیا ول حضرت ایت م شی ک بد یکا وشپدرواتن سے وس کے مطابق صرف یدک نا ند یدگ کی وھ ے؟ نے 
ححقرت غاب تکوطلاقی د ہی اح فر ایا تھا 
ٌ پاککرو سے نا کیا اجاز تکا ری 2 
قال إوَاذًا اسْمَادَتَهَا فمَكَم ا ضونگ قَھُرَ ادن لِقَركتههلیٰ الله عَلَیِ عت مل 
الک رْتْنْمَامَرُفِی تَفْييَ فان سَكَث فَقذ رَضیّث۱(4) وَلىٗ جَبَة السا 
رَاججَ ءِهَا تَسمَخیی عن إِظْھَارِ للا عن ار وَالطٌّك ال لی الرِْمَا 
مِن الشُگُوْت یخلافِ َا اذا بَكَٹِنَه كِليلُ السْحْط وَالْكَرَامََة .وَقیْل إِدًا صُجگت 
کكَالْمُسْمَهرنَهِيِمَا سَیعَث لا َكُوْنْ رِضَاء وَإذًا بَكت یلا صَوْتٍ مین رَڈًا ۰ 
رجمہ 





مصنف فرماتے ہیں :جب دلی ال سے اجازت ماگے'ادردہ امو رہے یا نس ےق ما جازت شار ہوگی۔ ا لگا 
وٹ بی اکر لی ار علیہ ےیل مکا ریف مان ہے :”نواری لی سے اس کے موا لے می متلو مکی جاف ےگا گر دہ خزاموش ر ہو 
راشیشار ہوگی'۔ ال وجہ ہہ ے: ا معال یش رضامندکی کے پہاوک تچ حائل ہو جال ہے کیونک دددگ یکا انہارکرنے 
سےاعیاءکرنی ہے کرت دید اک نے سے جاموکری ہے )اورٹس پ نا پاٹ رہ ےکی ہذہست ۃ یا ہ رض مند کی دل ہے۔ 
ال کے برخلاف اگردوردپڑےا میا خیٹی اورناپین یدگ کی دیل ہی ۔ ایک قول کے مطابق ارد وابیے سے یے دو اق ااری ْ 
اس کا جواکی ان ےکا ہے یہ بات رضا مندیشیازکن ہوگی اوراگر دو وا کے خی رروپڑ ےل ہہ بات مس تر کر شا ہیں ْ 
ہگ۔ 
شر 
(0) مرےمنمں ِ۰" لویل نے ارشاوفایاجوخافا نکوارین 
ہودہاپےٹس کی دی سے ذیادو تقر ہے (لڑنی من ) ہے ج ٹک ہنواری سے ا کا والداجازت حاص کر ے اود ال کی 
از ت اورتفوری ا سکا(۱ازت لیے وت ) امش رہنا ہے۔(سطنضسائی: جلددوم:عد مر 1177) 
(٣)حفرت‏ زا لکش یقہزشی ا رخنہا سے روایت س ےکحعفرت رسو لک ری ال علیہ لہ یلم نے ارشا وق می کنواری 


موی گا ہے 











[ فیو ضات رضویه (جلڈم) 
لکیوں ےان ےق فیھلءکر نے کے دقتدا نک اجازت حاص٥‏ لکرنا چا ہے لفن نسائی:جلدددم:حد ٹل 9)() 
عورتکا خودق رک نے می فق شاف یکاموقف 

حور تکاوٹی خدقہنکا کے :یا ا کی دوس ےھ کو ول ہنادے جوا لک خیاب تکر تے ہوئے کا عکمرے. کین 
کر پل ال علی یل مکافر مان ہے ': دی کے انی را نمی ہوا“ سن الوداودعد مشیر( 2085 ) 

اورائکن باچرنے ابد ہرد شی ان تھی عنیردای تکیا ہ ےک یکر مکی ال علیہ لم نے تر مایا :کوک عورت" یق 
عورت کا مکاح نکر ے؛اودضہ ای اگورت اپنا لاح خووکرے * : : 

حعافظ اہن پچ ررجم الہ میلو الرام "یٹ سکھصت ہیں :اس کے جال ثفات ہیں. اور ام شا اکرے خ8ش یر( 1/ 285 
) یا ےچ تراردیڑے۔ 

ایر اسلاسلام یں صنعائی کے ہیں :اس بی دی ہج ےکور تکواا کاخ وکرن می سکوئی ولا یت عاصس٦‏ یں 
اورندئیا می دورکیگور تک وی ےکا عاصل ے٠‏ ...چنا نت دددل ای اور ا ازت سے اا کاخ ا 
پلوروبیاوریلور کی لی دوس بی ور تکا میا بھی نی کر تی برعلا کاقول یی ہے۔ 

اورشانق کاب "نی المحتاج "سے : .-٭ 

( عورت اپنا فیا خودیہکرے ) لین دوس یھی حا جس نہق ا جازت کے ساتھ اورنہجی اخ راسیازت کے وو توواقیر 
داسل کے کا کیا لکل ب نما ءا ےا یجاب دقول برابر ہے ؟کیوکنشرم دسا واوراصل جم ال کے حدم میا نک نار دو ال 
رح کک کیامون مہ دا ٹیس ہیی اور ین کے لا یئ * 

ان باج نے زذای کیا ےکہ *: کوگ بھی عور تی دوس کور تکا لاح ص تہکرے اور ند جیورت انا اح خووککرے 
ا داٹنی نشھخی نکی ش زط رن سے روا تکیاے( ربغنی المحتاج ( 4 .([ 239 ) 

اں ابا رک سو سرت می فا ار یئ و لاغا مو متخ وارے 
اراس ںی جااب ےمقررکر ول رےے_  ٠<‏ 
وی کے و ای دوسرےکااجاز تا لیا 6 

ال طوَان کل هد عَبْررَلیٰ) یی اسَامَرَ ْر ال طازرََِخَيْرّة آزلی نگ 

طلغ رگن رِضّاعتی تلم یہ4 ضا السُکزت لِقلَة االْقاتِ الی کلایۂ قَلَمَقَمْ 

٥لألَةًعَلی‏ الرِصَا وآز وع کر معتَمل الا تا رو لاج ول اج فی مق 


ج مر 


غَیْر ال زایا ء پوتلاف تَا يک گا الْمسَأمررَمْول الولِی نَم تام ء وَبتَرُفِی ۱ 























9ا 


الاسْْنمَار سی الزوُج عَلٰی وَجُو تق یہ الْمَعِفَة لتطْهَرَرَعْمَهَا ِنه مِن رَعُيهَا عَنُ 


تصاحب ہدرای نے فر بابااوداگروٹی کے علادوکوگی اورائیاکررےلششقی ب وی کے علاو: کی دوسراال سے شی معلو مکرے پا 
ایاو لی( می لو کرے )جس سے زیادوق ری ۶ز سو جودہو( ]شی دوولی دورکاعزی: ہو )لو رج گارشا مندریی اس وقت یل 
یں ہوگی جب تک و وکلا مک کے (رضا مدکی ظا ہر نکرے )ا کی وجہ ہے ہے :موی ائ رہش کےکظا مک طر فک نکی 
وج سے دی ہوک ہے ضا ند پ دلال تی کر ےگ اوراگرکریھی د ے تام احمال ایا ےگا۔ اہ کی مان 
خاموگی کب اکنا وضرور کی ردرے ہوتا ےاورولی کے عل وخ کے يیے ا یکوئی ضرور کیل ہے جک انس کے برخلاف 
صورت ہہ ہے :جب دل یکا پغامرساں میراجاز تطل بک رے( لف ہوگا دو لکا قائ مقام ہوگا۔ 
اجازت لے ہو ےش ہرک نام لیا الع رع سےممت رہوگا جن کے ذر یچ ان کی لن ہد جا تاکسا کور تکی اہنس 
میں رقبت یا ےرت دا اش ہو جائۓ۔ ٹیا کے وقت رکا کرک ناش یں ے 
خاموتی میس اظہار رض مندگ وک ی کے ساتھ خائ ہے 
ححفرت الو پر ہکیتے ہی ںکہرسو لکریگمص٥لی‏ ال حیسم نے فرباا با ہکنواری کورت سےا 7۰ کے بارے مس 
اجازت حاص٥‏ لکی جاے اوراگر ووطلب !جات کے وقت ما مو ر ےتال کی خاموٹی جیا ا لک اجازت ہے او راگ رووا کارگر 
د تو ال پ بج کیا جاۓ (ت ری الوداؤد ہا ل) دای نے ال روا تگزتضرت الو موی ےأف١‏ لکیاہے_ 
شمادی با ہکا معا لہ اضسالی زندگ یکا بڑااہ موڑ ہوا ہے اس موڑ پر زوش نکی شی وخواشس ےکی لغم الد مین اور وی و 
سررس تک ابی فیملہاوراس می اد در کیکوتاعی اور ردأشمندی ذ شی نک پورگ زن رکنم تاد تی ہے۔ اس لے ش لیت 
نے ہر ہا مسلرا نکوخواومردہو یاثدرت بی دیا ےکردہ انل ھرحعلہ پر اپنی مرشی وخوا شس اوراپی پیندونا ین دکاپوداپبرااظہار 
کرے۔ ای عو پہگودقوں کے باارے ٹیل ال کے ماں اپ اود و لی صرپرست بیذیاددزوددہاگیا رووا محاطرش اپ 
ذالپندراپندیکردارتراردد گی گور تکوخو دی سذ ہن یھٹکا موق دی اور لک ا جات دمیشی بیکوئصل فی ہبکھیں_ 
را کی اجاذت کے پاادے مس مآ سال بھی دی ےکا اک رکوئی ورتیشرم د کی بج ے اپتی جات دم رش یکا زبان ے 
اظھائی سک یق ا کی خا موی یکو کی ا باز تمچھاجاے- 
لن یہ بات ذ ین لی ر ےکور تکی امش یکو کی اجاز تک َائم مقام ہوا صرف ام کے ولی کات میس سے لشؤ 
عورت اگ راپ و یکیطلب اجازت کے موقح پر امیر ہےتذ ا کی خامونی ا کی اجاز ت تھی جا ےگ اوداکروٹی کےعلاد 
کون اوراجاز ت طط بک ےق ئل صورت می کورت کے _لۓ ضردری ہو دہز ہان ےاجاز تددے۔- 





فیرضات زضویه (مٹم) 

کنواری دید ہک اجازت کے نی رفا کر نے یل ناہ بنقماء ۰ 
حعفرت ال ہریرہ سے ددایت ہ ےک سول ان صلی اٹ علیہ دہ یلم نےفر ما کہکنواری اور ید د دوفو کا تکاح ا نک ا جات 

کے یی ہکیاجاے او زکنارگلٹر یک اجازت ا کاخ مشیر ہناے۔ اس جاب میس محضررتگم راب عائ؛ عا شور مک ناگمیجرہ 
ہے بھی مردیی ہے۔ خر ال مدکی حد یٹ نک ہے ای برا لٹ مکائل ہجےکہبیدہکا کا ا لک ا جات کے بش رتہکیاجاۓے 
اکر چراںکا واللدتی ا کا شا حکرن چا اوراگراس کے والد نے ائ کی رضا مندی کےاقی شیا حکردیان اکٹ اب یلم کےفزدیک 
زیاح ٹوٹ جات ۓاج بکیکنوای کی کے مکاح کےٹتللق علا رکا اشتلاف ہےاکٹعلاءکوف اوردوسرےلوکوں کےفزد یک اکر پالقہ 
کنواری لک یکا لیا ا باپپ نے ال لک رضامندکی کے اض کیا تق رئیا ٹوٹ جا ےگا لا ءید بین کچ ہی ںکندا رکیل ڑکا 
پاپ گرا لکا نگا نکر دے تو ا لکی عدم در ضاکے بادجود لاح چائز ہے امام مالک ین الس ء ش اتی ء اد ال٠‏ ہکا موی 

ہے۔(جات تک ؛ل الد یٹ )٢۷‏ 





ححفرت عا تفر ماتی ہی ںکہرسول ارپین نے فر مایا اجس مور ت کا نیا دی شک رای ہوق ا کا نیا باٹل ہے ان کا ماع * 


ال ہے اگرمردنے اس ےصح تک رق اےا وج سے مب رلےگاوراوگوں یں ہن ہو ا دشاذولی ہے ا کا جم کاکوگی و نہ 
ہو۔(سفناابن ماژہ: جلددیم :حدی ٹیم 36) 
.زکرم کے عد شرط ہو کامیان 


ہپ ولانشترط تسمَة المَ٦ر‏ مو الصٌحخ لن اليگاع صَحِيْح دنہ َو رَوَجَها ۱ 


الو فسَكنَث قھُو لی مَا٥َكرتَالن‏ وَجْة اللالَ فی الکو لا َخْتل تم 
خرن ا ُسْرْ بن فی اڈ از الله يِٰة ای عَیقة رَمۂ الله يف لهّعاء 

وَلوْ ان رَسُولا لا يُشْمَرَطٌ اجْمَاعًا ول نَظَایر 

تر 

وین روایت کے مطا بت مہرکوذک رک ےکی ش میس لگائی جات ےگ یکیونگ اح اس کے یھی درست ہوتا ہے .کر ولی ای 

لک کی شا کرد ہاور جب اس لڑک یکو ہیاط تی ےتذدہ امش رات ےو ا ںکادج یکم ہوگا جو ہم پیل کرک گے ہیں 
الایدڑےے لکوت یں ولا کی دنن یں ہول یراطع د ہے والیخ گر فضولی* تاس مل عردباعدالتشرط 


کوگی ۔ریاام ضیف ینز کیک ہے بیلص انی حعقرا کی راے ا کے برخلاف ہے رلک ناگمردہ ام سال ق ال بات ' 


اتی ہے یشریڈس ہوگی اور سک اترم جودہیں- ‏ 

















فیرضات رضویه (طثٌ) ۸ھ 
عہرذکرنکرنے مرنفی خر اہ بکابیان 
حھضرتے ماقم تن اہن" دکے بپارے میأئ لکرتے ہی ںکان سے یکن کے اتی پ ھا گیا فنسح نے یں 
عورت سے کا ںکیااورا کا 77 مر رک سکیا او کر ال نا“ نے ایی خول ئا کیاتھا ایی ابی بوگیاکےساتھجما عکیاتھااورزر 
خلو ت یہو تی ۔ک را سکااتقال ہوکیاححفرت این سور نے ا ایک ہی تک اس مل فو دینرکیااددیچلراپنے اجتچادک جار 
خر کہا حور تکود ہم ر ےگا جوا کے ادا نکی گورتو ںکاے( یی انی کی مد ٹکو ردیاجاونا) شا موک ود 
ای اودالحورت پش ہرکی وفا تک عرت؟ بھی داجب ہو اور ںکوغی را بھی ل ےکی ۔ یک نکرتطرت' تمعقل بن سان اگ 
. کنٹڑے ہوئے او کے گ ےکن کی سکیا علی ہویم نے ہار ے ادا نکی ایک حورت بردرم بنت داش کے پارے نیس کی 
مم دیاتھا جوا وت آ پ نے بیا نکیا ےرت ان سعودیہ با تدنگر بہت نیٹ ہوے۔ 
۱ (تر ری ایودا و وشسائی داریی کو7 شریف: جلارسوم :حد یٹلم 409) 
ححضرت این سسمودکوادث قحال یٰ نے ےلم نل ذ رات دذکاوت اودد مم وف راس تک دوات ہی فراوالی کے سا تیر عطا را 
تی بھی ایھ ہن ے نیا بی بے پناقوتۃ اجناد کے ذ رمع ال رع مل فر ماد پیتے تھےک ردق رن وعد یٹ کے پل مطالق 
بہوتاانہوں نے انی قوت اتاد سے ا کانثرتی فیعلہ نایا ایک عھالی حضرتمتقل نےعل الاعطان بی شہادت دک تضرت ان 
سحودکاہرفیم لہ یکم مل او عل یلم کیم کےئین مطای ہ کون یکری مس ال علہ ریلم نے ہنی اہ یتم کے ایک معامد 
می الیاجی ڈیصلہصاددف مایا تھا چنا نی حضرت این مسعودنے اپ ا بات پ بت ذیادوفوٹ یکاانارفر مکی تھالی نے مر 
رہ برک مائی درم را فیل نکر لی اوف علیہ دیلم کےعھم کے مطا اق ہوا کور الا متلی رم تی او سا کی ایک بماعت 
کا ینک تاک ہا خوزت می کورت حدم دنو لک وج ےہر لق دارل +دلٰ ہال ال پعدت داجب لَّ اد دا وہر 
کی میراٹ یج لق ٤ے۔‏ 
اس ارے می حضرت امام شاأقی کے دوقول ہیں1 ای تحت کی کے موافی ہے اوردد راقو ل حضرت این سعودکےطالق 
ہےتحضریت امام نم ال ضیف او رحرت اما ما مالک ودی ہے جوترت اہن سحودنے میا نک سب 
مر ےکچ ں؟ ہش کورت کےا رات ہیں جوا کے پاپ کے ادا نیناوق کا ان اتوس شش 
اس کٹل ہوںظر الپ ءز مانرکشل ء یبدا ءپکارت دش بت لم وادب اود خلاقی وعادات تی - 
...ا لی خقلض نات مج سکی مال جس ہہ بات بیا نکی جانک ہی ےکوگ ینف س یکو کیل مقر رک ےو دد ول 
مر رکرنے وھ کیل کے پاس اہ ےکی پا یسا ںکوی کر می کی :یں سی معنرد لکررہاہوں وی رق امام وی علیہ 
رع کےےنز دک ایی عصورت می تنداد ا عدالت شر ہوگی اوراس کے بضیراطدام میس ہہوگی جیص ان : کے فیک ایی 
کوئ چزش ریس کی اوراطلا عمج رہوگی۔ 








فیوضات رضویه (ل٣م) ‏ زا 


یرتمک رن کامیات 


سر ور 








ور اسْتاقَنَ دن ِسَاا ز4 زلم لی الله عَليه لم اب 
ُنَاوَنغە(۱) وَلَيَ السظْقَلَا یذ عیب وَقلَ الْعََاءُبالْسمَارَسَةقل ماع ہ ِن اي 
مم 


“گک(د )یر ےاہازٹ گا ہے قوذ ا سکی رضامندییکولفشی ا کہا رضردری ہے۔ ان کی مل بی اکر اضع :م۷ 
میفرمان ے: خی فدرت سے مور وکیا جا ےگا“ ال لک وہ ہے: :شی بثودرت کےتی می لابا تکرنا عیب شا کی لکیا جا تا درا ۱ 
میس( شی شدو نکی کات تج ہن ےگا وجہ سے ) حا مک یکیفیت لف وی ےت انی کے بارے میں با تکر نے مکی 
چز انیس ہوگی۔ 

)١(‏ اغص رج الحارثی فی "المشند“ من حدیث ابی ھریرۃ رضی الله عنہ: "لا تنکح الثیب حتی تشاور“ کا 
فی تعلیقات العلامة الحافظ قاسم بن قطلوبغا علی ”الدرایة“ : 
ا نکی رضا مندی تلق احادیٹ 

()حفرت عد قکندی اپ والد سے روا تکرتے ہی ںکبرصول اھ نے فیا اٹیخوداپنی مرش یکااظمارکرےاور 
کوار یکی رض مندی ما موی ہے لسن این با جہ :جلردوم:حدیمشن مر 28) 

(۲) حفرت اہن عباس سے ردامت ےد ای ککناریلڑکی نیل کی خدمت میں حاض ہوک اون لک یاکہال کے والد 
نے ز یق اس کا جیا حکرادیا ای نے الک یکواخیارد یا( سن این ماج :بلرریم حدیٹ31) 

() ع ہدالتین بن زی اورٗی جن بیز ید دوفو انارک ہیں دروای ت کرت ہی ںکران مل ایس غخدا نمی نے اپ نٹ یکا 
نیا کر دیا۔ بن یکو با پکا ینا پیند نآ یاوواڈز کے رسو لیڈ دی خدمت می نحاض وی اود یہ بات گن روآ پ نے باپ 
کےا عکوروفر ادا چا نے ابلا جن الم رس لاح کیا صحفرت کی بن سعیرفریات ہی ںکہ مکی شی (مطلق یا وہ 
.یں سن این ماب :جلددوم:حد ینم 29) 

()حفرت ابد ہریرہ سے ردایت ےکپ ھن فر مایا یکا کا کرای جاے یا لت ک کا سے اجازت ل جاے 
اورکنواریۂکاٹبھی شیاح تد کیا جاۓے یہا ںت کہا سےاعاز تل جا اورکنوار یکا خا مو رہنااجازت ہے 

(ستن وین اہ جلددم :حدیٹنم 27) 

(ھ) صقرت ابی عاس فر مات ہی ںکرسول ایل نے فر مایا شو ہروا کورنت ( وید دیامطاقہ ) اپ وٹ ےزیادەاپے 











فیرضات رضویه (طہم)ْ 
شوقن ری ہے۔ اورکنواری سے اس کے بارے یش اجازت لی جاش گی نے عونت کیا اے الد کے دسو لکنواری ات 
کرنے سے شرمائی ہے فر ما ا لک خام شید ہنای ا لک اجاڑت ہے ۔( مع این ماجہ: جلددم:عد ینہ 26) 
علام لا الج نکی شیع الر کھت ؤں- 
کرلک کوفکا کی اطلاغ یذ نیا رکردیا نچ ربعد می ان ےکہائس داش ہوں :پیل ددشدہ ناج ال سے اکن ہوگا 
کیکدوا اکن ےکا وج سے انل ہو کا ہے۔ای وہ ےنتہاءکرام نے فر میا کالمیاصورت می بت”تی کے وقت دوبار اح 
کنا پت رہوگ کیونک ہا اجک ناج اک نف تکاا ہار ہوتا ہے(اس لیے پہلا انا نر تک وجرے ہوا۔ 


سے ہہ" 


(دفقا کاب الگا راب ال ل۷ 

وٴاودیا ُنعورت 00( مرا ہپ ازلدہ 

ول اور عاتل الع عورت کے ہیا کے جاب شی انقیار کے ھوانے سکاب وسنت کلف ولا لکی رشن مم رفتی 
اہب پافحیل صبز بک ے: 

رت اما یبای ورام او یف کے ایک قول کے ماق عا لہ بالضثورت کے لے ولا یت شر ت غیت ےے۔ 
2اس انی ء ال انا ) 

اس سےمعلوم ہوا کہ ولا یت شرکگت کے مطا ای عا لہ ال ہکی رضاکے مزاتھد وی اجازت ض رود ہے۔اما این زم نے 
بھی لن می بجی موتف انی رکیاے۔ 

جخرت امام ابوحضیفہ کے مطائی عا لہ بلک شیا ا لکی رضا سے مضعقد ہو جاجا ہے لگر چہ وا نے ا کا حق لکائ نکیا 
پو۔(سرغیسنانی ہ الہدایة ) ابام!اوضیفہ کے نز دک ال یصورت مر اثورت پرلازم ےککنو( ما شی جوانے سے ساوگو 
ماگی ) میں نیا حککرے۔اگر دو یروٹس نیا کر ے تو کا ول ا کوامام وت کے پا لے جا ے تو دوان کے بای تفر بی 
کرادےگا۔((اما کاب الا جار ) سوا یل ایک ہدنک توازن ہےکرددگورت اپ ہم پل دای آ دی ے نیا ںکرے 
گی .فور تکون فا لیے کے باوجوداس کے لیے و یکوا خی رثکا د ینا مت ہے۔ا ما شائی کے مطا تق عورت کے لے اپنامعائل 
این وٹ نویس کر امس تب اکا گور تک طرف بے میا یکیفبدت نہک جاگے۔ 

عفرا ت جا بلہہ شا ہاور مالکیہ کے نز د یک عا فلہ جال کی اجازت کے لخیرا نکا نیا ںکر کت ہ کرو وکنویں کا حکرنے 
اد ہیں _نیرکنومںؤاح ٤کرنے‏ پہثدرت یا دنگراولیا رن کا کااختیار ہے .(امضنی :مز ب ؛ بای ا 

دی کےاس افقیار کے باوجودکورت سے احجازت لین کے ستجب ہونے مک یکوا تا نیل ہ ےکس یل دلو ںکوشہات 
سے پا ککرنے او را ختلاف دورکرنےکاسبب ہے ۔( این ق رام ہءامفنی ) 











فیوضات رضویه (ملثم) (4۳۷ تشریحات ھدايه 
سی دوس ری وج سے بکارت زگ ہون ےک 2 
راڈ زائٹ بَکارت لوا عَيصَواز راع از تٹییس قَهیَفِیْمُکُم الانگار) 


0 ص ص ص7>-“ٹ 7+ ع>‪ +91 
لن بِکُر عَفیقَةلن مُصٍيَھا اَل یب لھا وَمنۂ الب كورَةوَالْكْرَهوَلنهَا تَسْتَحبی 





لِعَتم الْممَارَسَة طوَلز زَالٰ بَگارَتُهَا طبزنا ھی كُذْلِكَ عِنْد ابی ۶ 

اڈ لھا وه مه وَالْعَابةرَلكَوِیبْ ٠‏ ۱ 

َبیٰ عَیْقةاٌَ الا عَرَفُرھا ِکرا لها اي تعن ليکُکی سکیا 

تر اھر عَیِْث عَلَق یہ آخگاا: آگا ال قد تيب إالی مَْرہء تی لَز هر 

عَالْھَا لا يكُتٰی يمُکُویهَا ٠‏ 
تم 
ودج بککاگورتگا پکارت ال ےکی وج ے یا یف کی وج سے یانٹ مکی وجہ ے یا زیاد درو چان کی وجہ سے زال ہو 
جائےتذدہ اکر کےگم یں ہوگ کیونک و تقیقت کے انتبار سے باکر ٤ج‏ ہے ۔اا لک وجہیہ ہے :اس کے ساتمحب تکمر نے والا 
سس کے ساتحوصحبس تکر نے والا ہلا فردہوگا۔اوراکی سے لف اود ماخوذ ہے (جو لم کے یلپ لکرکچ ہیں )اوران 
مخز ہے(جوں کت ہیں )ا کی ول بیھی ہے:و ہمد مارست'' عو مارش تک و سے ج اکر ےگا اک ری 
لک یکی پکارت زنا ءکی وج ے زال ہوفی وق امام الولیفہ کے ند یک ا ںکائ یع ہوا ۔امامالولیس اما مگ رادلام ش لیے 

فرمات ہیں:اسی صورت یں ا کی ماموٹی راکنا لکیا جا ےکا کیک دوعقیشت کے انقبار سے شیب ہے کیوکہای کے 

سات معب تکرنے وا لیٹس ل(ریگ لکرنے والام دوسا رد ہوا اورائی سے افظ او ماشو ہے (ججزاءکو کچ ہیں ادرافظ 
الڈاب(لیٹ/آ ن کیہ )او یھو بت( دوسرکی مربراعلا نک/ر ا ماخوذہیں- 

امام ائوحفیڈہکی دیلل بیرے :لوگ اس ےکنوار ا یک ہیںا وہای کے باتک ن کی وعرے ا بتقیرکر یی گے ال 
وج سے وولڑکی ا ے از رہ ےگا انل لیے ا سکی موی بر اکتفا وکیا جا ۓےگا اکس وجہ سے اکا سے میں مل نہ ہو 
جاک ۔ااس کے برخلاف جب شیک وج سےا نیا فا سدکی وہ سےا کے تموعحب تک گنی ہو(ن ملف ہوگا ا سک بج 
یہ ہے :ش رایت نے اس با تکو ظا ہرگردیا ہےاورائ سے اکا تح کیا ہے لکن جہاںکک ز :امت بے تو ا لک بردہ تی 





وسے.۔___'' _ 










فیوضات رضویه (ہلٹ) 
سب بے یہاںک کک گرا فور تکی عالمتمشبورہوجاۓ لم[ اگرووبدنا مقورت و ) ا کی امو یکا نہیں ہوگی۔ 


مم 

ای لک ارد و کارت اپ ےکی وج اش آن ےکا وب ے ساٹ مکی دباع رزیاد هد ان ےکی ہے 
پٹ جانا ہے ووکورت اکر و شر ہوگی کوک اتی عقیقت کے اتقبار سے دہ پاکرو تی ہے کیوککہ اس کے ساتمونحیت 
کرنے داش دو پپگٹس ہوگاجواس کے او کر ےکا .می ویجرے 71+ 

یہ لکوککتے ہیںاورنغ ناحجر 'ماشوذ جو کو کے ہیں۔ 

ا لئے امک اثورت سے اجازت لیے ہوئے'ا لک خاموقی ا لک رضا مندکی شا ری جا ےگ سا بک ٘ب ے:ا لکا 
مردوں کے سا تتل یں ر انس کے نینج مم دہ رض مندکی اہ رکرتے ہو ےش ماجال ۓگی لیکن ایا کید کارتز؟ 
کی وع سے زال ہوجاتا ےدام ینہ کےزر یک دہ اکر دی شار ہو ۔امامابولیسف اما مگداوداما شا نیا نے ىی بات مان 
گے :جیورت ںا کی خاسوٹی راکنا کیا جا ےگا یک ہد وا تقیقت کے اقار سے یہو گی کہا 
کے رحب تکرنے دلٹل اس کے ایح تےکرنے دلا ہیں ہوگا۔ 

لف شی ےضتعلق ایک لوت تو ےشن ی1 غرت میس سے والاظذ اب ای سے لفط ا با خوذ ہیی لوٹ ےکی ای 
سےافظ و یب گا خوذےجودہ رک مرح کن نے دانےالاناہاا تاس لے چا کے ساوح تکرنے ولا ۱ 
مٹس در ٹس ما وا بھی کی قراردیا جا گا۔ 

امامالوحفیفہنے بر دیل جن کی ہے :لوک اسےننواک ری کےطو رن جی جات ہیل نی کرو کےطو یہی جات ہیں۔ 
اں لم اکردہ او نگیو چڑا ای کین ایب شارکی جا گار یخوف ای کے لے بو لی میں رکاوف ہب الا سک 
خاسوٹی پر اکنا کیا جا ےگا ہکرس کےم ئل دہوہاے_ 

انل پہائت ان کیا جاسکا ہے :اگ کی کے ساتحوش ہک و ےےافاسدلا کے :تج مم صحب تک بای ون اس سے 
بارے مآ پ بک میںا:دہشیہجیشارہولی ہے اوراس کے لی رضا مدکی ضردری بوثی ے ۔رمصفف نے ال لکی وج یر 
میا نکٰے: ذش اعت نے ال کی دی تکونھا ہرکردیا ہے۔ اس ک تلق احکام جن سے ہی اور وہ ا کا ہوا ے کرای 
کے نیچ می اس بعد تک ا دای لا مہ چالی ہے اورانل ےن مہنا ہت ہد ہے وٹیرہں 

ین یز کے معا مس پردہ اتی ضردرئی ہے لئے وہل ا کا خا مق یھی رضامندکی شارکی جا ےگ یلین اگر 
ا لکی حالتہشتمر:دجاۓ ن[نی دوبدناممکرت +ؤتذ ا یکی خامٹیکا نیس ہہوگی نشی رضا مندی یکا ہا رضروری ہوگا_ 








فیوضات رضویه (مغم) ۳۳ 


شیا کے بارے می ںکورت ومزد می اخلا فکامیان 
وذ تال الرَريبَلَفَك الام فَسَكتٍ وَقالّتْ لَّتْ رَدَذُ 
رَحَۂ الله :الْقَوْل قَوْلء ون الشُکُزْت آَصْلُ وَالرَةً عَارِ ض ء فَصَارَ کَالْمَشرُوط 
اوضاز ئی (ازلة نیپ لناد. رََخْ َزلَِ بای زازتعا كَ 
الع زَلْمَرنهُتَذتَفۂ اك تْكرَة ء الو وع یڈ می رڈ لَديقَةء بجلا 

ذ ایا یی ا رکز وج جا ہر تل 
رع بت الگا خ ال تر مغوَۂ اعم , ون لم نکنل 8+ 1 
عق رن اللْۂ هی تَة لانیتلاف فی اَفْیَاءِ اليّة متاتاكقی 





الاَغرّی إِنْ مَاء اللَهُتََالی 
مہ : 
ایرپ( نی متمرے کے دوران )شوہ ری کے ہیں جب اح کی اطلام ای تم خمامزش ریئیس اورگدرت ہے کی 
میں نے ؛ سےمستزروکردیاھا" اس پارے می عور تکاقو لمت رہوگا ۔امام زفرفرمات ہیں: :اس پارے میں مردکاقول مت رہوگا' 
سی ناس پل ہدقی اترک ن ایک مارض ہے از ا سود ےکیطرع ہٹس یس (سودش مکرنے کے انارک 
شرطموجدہواور پٹ بر تگزرچانے کے بحدائس سودےکوروکر نے کا وو کرے۔ ہم کپچ ہیں :مرد دلو کرد ےک قد 
ازم ہو کا سے اوراب ددرت کے سساھحبتکر نے کا ا لک ہے ییکورت اس بات کا گار ارکرری ہے بیگورت انارک نے 
ول شر ہوگی اور کی خالل ا یش کی رح ہوگی: جس کے پا لکوئی ودیت رش یکئی ہوجب وہر ڈو یکر ےک ددود اعت دائل 
مر چا سے لکن ای رکا ملاس کے بخلاف ہے نہ لا ہو نا اعد تگزرنے کے ساتھھ ظا ہرہو کا ہے۔اکرشوہرگورت کے 
امو رٹ کا شھوت پٹ کرد ےو مکاح لازم ہو جا ےگا کیک ا نے اچے وو یکاشجوت شی کردا ناک رمردکے پا ا 
کو خوت ز وق عورت بن اٹھ لا نیس ہوگامیاامالوعنیفہ کن دیک ہے۔اود یچ یں کے بارے میں حلف اٹھان ےکا 
مزلہ ہے چوتتق کاب لوگ یس1 ےگااکرانڈتھالی نے ا م۔ 
ازکارگور تکومستل رود معت پر تا لک نےکایالنا. 

علامہعلا لن فی علی ال رح کھت ہیں -ا گر مابپک نے موۃرعسےکہاددنعت وائی لکردو اس نے اکا کرد اتا مرے 
ال ودلیت تی ہینویس اوس کو جا ای دہاں سے دہضری یت لکردیاحالاک دبا پا ںکوئی ایا یٹ تی جا بے ٠‏ 














فیوضات ر ضویه (جلشْم) 
یرام بیش+ کا پیت بل جا ۓ گا ت ودای کین لگا اورا ار کے بعد دیج تکوحاض رج یی کا او أ کا را نکارخود ال 
سے ہوا گے بعدود یت کا تر ارکیا تا ب تی ضا من ہے اوداگر یو یکرت ہےکرد ہت تم نے یھ ہبرکر دای ا نے خر ید لی 
ال کے بعدددایتکا اق ارکیا و ضا کیم رپااوراگ مالک نے ودعت وا کن ماگ ی شرف أ سکاخال و ھا ےکک مات 
ہے اک نے انکارکردیاکہیرے پا ود یی گی ہے پل اتارک ان یں ۔اوداگ را کوداں ےش نو سکیاجنب 
یھی ضا نیس اور دا ںکوکی ایا تھایس سے انی اس وج ے اڈیارکردیا ضا نی او گرا کا کے بعد پچ ہگوعاضرکریا 
کہ با انگ نے سک تھامکنڑیں لی ہدد اکا اپتے گی پائل رکھوق ی جدیدایدارغ ے اورضا نل او مالک کے سوادوصرے 
لکول سے اڈیارکیاے ج بی ضا می ۔ ددلیت سے مو ران ا ارکردیاشن بیکہاکبیرے پا ناریا ددلیجت ٹل ے 
ا بعدیہ دو یکر تا جک ےھ رک دد یت دای لک دئ نی ورس ہروا قائم سے بوگواہنتبول ہإں- 
(درختا رءکتاب الودیچ ) 
طاظام الین تئیعلہال جم کھت ہیں۔ 
موقر نے ددیعت اپ عورتکودیدی اور مرگیا و عورت سے مطالبہہدگا اگ رکور تبقی ہے چوک ہی یا ضا لگ تم 
کے ساتھگور تک بات مجر ہے اور کا مطال راب سی سے نز ہدگا او اکر رت ہق ےش نے منے سے پیش کودلیں ٠‏ 
د دای تا کی بات ھت ہے اوزکور تکوش ہرس ج پوت ہک ہلا ہے مم سے ود تکا اون لا جا ےگا 
(عا مکی تاب الوریت) ۱ 
چم کے ہیں مرکودہ پا کے مل وہ عق کے لازم پونے اوریشمخ کی مکی تکا ذکوٹ یکرر اہی ے جچی ارت ا ںکا 
انارکردی ہے نز ا نکی مشالل ار ہو جا گی :یی دن ہوتا ے شیا کے پا لکوکی مات کےطور بر رکھوائی 
گقہوادردو ہے سک :ٹس ا اماخ ت کردا ںکر چک ہو تذ این کاقول مع رہوگ 
امام زفرنے اس صورت عا لکوسودے یں انققیار رق سکیا تو ال کا جواب دیے ہوئۓ مصنف مہ بات بیا نکر تے میں : 
ایا نے می فوخ تکنندءکاقو لاس لے مع ر ہ ینگ ا ںکاقو لاہ رک موا فی ہے۔ائ وج سے تریس ہدوت کادکوی 
دار ہے۔ائ کیا دی اخ تارکی ٹے شد مد تگرنے کے بعزیہ بات ے ہو جال ےگ ک یش ہو گے اورفقرلازم ہو 
چکاےے۔ 7 
این ےکی ایک ذ بی صصورت بر :ا :اک رشھ راپ ڈو یکاشموت ڈی کرد یا ےش اس باتک مو تکہجب کور ےکراح 
ایدو خاش رد وی سی صورت م شو ری باتۂعت رہگ ا کیگیجودرت کے پا کوک وت کی ہے_ 
کرش ہرفوت پیٹ ینکر ہام اصول یہ ہے :جس کےخلاف دلو کیا جا دوانکارکرتاےاو نم اٹھا تا ہے-اب یہاان 
شڈ ای کر کرادت سخ کاب ہل ہکیائور تم اٹھانے کے ل ےکا جا ہےگا؟ مصفف نے یہ بات 





خر 





فیورضات رضویه (جہم) 
یا نکی ہے :ام لعطیفہک ےناد یک ال صورت مم رثودت ےم لی چا ےگی۔اس کے بعد مصنف نے می بات حا نکیا 
چرامورا بی میں جن ئن مدگ علیر ےکم مکی ان کے ار ےش اختلاف پایا جانا ےج سک دضاح تا مکتاب الد 
می کرییگے۔ 
لغ ھ کے پاٹ کیک کا جب دو کراۓے 
( ون وژ ناخ اللصَْیرِوَالطّؤيرَة نا ورََهُمَ الوَلِی بکڑا انث الصَیيرَهازَكَا 
زی رصم يك رَعة اي فی کر آاب .ِرس حِمَة الله 
فی کَیْرٍ الاب وَالْجڈ ء وَفی الب الصَفيرَِايَسَا .َء قزلِ ماب آقّ ال 1 لی 
اکب با غتارِ الَاجمو وَا ام منَرلالْمقام القَهوَةء لا اك وَِابَة اب تم نَم : 
رز ا ھا فا بے اکا پر رت 
النگاخ و بَتَسَعىْ الْمَصَالِع ولا تتَوَکَر لا بج المُتگا ن عَادَة ولب تق لت ء فی کل 
رتچ :لا رای عالشنِ عو گت وَجْه فو ٰ5 کرک 
بَاَفْوٍیضِ إئی عَمْر الپ وَاْجَڈ لفسُورِ فَققَيه وَبُمو قرَاتیه وَلهَذا لا يَمْلِكِ 
حون د2 ساس وت ھنو سی روا 








یڈ لی الک گا فی اب وَالْجة ء ء وَمَا فی مِنْ القُصُورِ اَظهَرنَه فی 
سَلپ ِلانَة الم ء ء بختلافِ التصَرّفِ فی المَالِفَإ و 





َإنَهََگرَر فلا یمن تَدارُّفُ الْعَللِ 
لئے اْرِلامة را شلرِمة وَتَم افو رلاتَمّے ولا لام وَجۂ گزلہ فی لْمسآلا 
الشَايَة ا اباب لئدڈوثٍ الرّاُی لِوُجُود المُمَارَسَةفَاک رت الْحکُم عَلَيْهَا تیر 
وت ما ەَگون ین تَعقُّي لاجد وَزرر َء زا مُتَارَمةَُخَدک الا یڈون 
الفُهَْوَوَقَيْةاز الحُْكُمْ علی الضغَوء دی زی کات یت ره صلی ال 

لی وَسَلم بالگ غ إئی ات6 بِنْعَبْر َصْلِوَالْرَیبُ فی اتصبَاتِ فی وا 


درو 


النگاج کَالَرِیپ فی اْإرْثِ وَلَبَة تَحَجُوْبياكقَرَبِ . 








0 


چس._.___'_' مم 








فیرضات رضویه(بلٹم) 


ا 
ناپاغ ‏ کےاورناباغ لک یکا نیا حکرد یا جائز ہے چان دوفو لک شمادی وین ےکی ہو خواودولڑکی جو نبا ہے دد اکر 
بل باتیب لو نلیا کا ععب ہو پاپ کےعلادولادگراولیا کے پارے مش )ام کک دا !ملف بے جم پاپ 
اوروادا کے علاوو 2 وگراولیا کے بارے میس )ام شاف یکی را ہم لف ہے۔ ای رح اس نا با گی کے بارے می بھی 
اخلافٹے ویپ 
امام مالککی راےکی بے ے:آ آ زاگورت پ ولا متضرورت کےاعتبارے موی ےاور یہاں دوضرور تل ے 
کیونکنابالغ مر یی پال اتمم اپ کادلا رکز ے بت چا درا سکخلاف لوس لہس 
کےمطاق ےکی دی ہیں )او رکیونکہ با پک یک دادائیس وکنااس لے اسے اس کے س ات شا لئ کیا جا ےگا- 
ھم رکچ ہیں :انیس ہے ہمہ یقاس کے ہطاقی ہے کوک حا ختلف مداغونضکن ہوتا ہے اور یماخ اس وتت 
یی لے ہیں جب دوںطر فک لبرہ ڑھام روا بی ےلکن پرز مان ی سکنو تا ریس ہوا سی ےب نے 
ابا ون ےکی حالت شی ولا ی تک برقراررکھا تاکہرد کوک تطاظتکر گے ۔ ا شا کےقو لک وہہ ہے :باپ داداکےعلاوہ 
کی اورکو یمعاط ہپ ردکرنے سے نظ رکم نی ہوئی ینان کےعلادہ جو دیگررشے دا ہیں ا نکی شذ شقت م کی پل بل 
ہے اور مضت دای دودگی ہوٹی ہے ۔ می وجہ ہے :الیادورکا دی مالل یتر فکرنےکا ماک نی ہوتا۔ ھا لاہ مال یا می تک 
ہے و اسے ذات ٹیل تر فکر نے کا لک کبھیئیل ہون چاہے جو برتراوراہم میڈ یت مصتی سے مارک دیل مد : رت داری 
می شفقت پداکرلی ۓ جیا کہ باپاودادائش ہولی ال تال مم کی اگ ال ےم اے لا یت الام ۂس بک کےظاہر 
یرد سے ہیں چیہ مال یں تصر فک رن ےکا لف ے کین راس میں گراربایاجا نا ےو ا تک لکاب ر۱ یں ےی 
لیو راس وتی ولا یت نا ندودرےگی ولا زمکرنے دای ہواو رتو ر کے ہم راوولا بیتالنرامنا کیل ہولی ۔وومر۔ ے کے یں ان 
(ام ٹا ای )گی را ےکی وہ ہے ہگ یکا یہنا اس یل رائ ےکی تید یکاباعث واکرتا ہے کیوکہاے از ددای زمدگی سے 
ایت حالیل دی ہولی ہے ال لیے اس کہم او رترب ےکا خیال رھت ہدئے ا کے بارے میس بی فیصلہ با ہاے گ٣‏ اہ 
آسائرے ہما دیل دی ے: جم پیک رکر ہے ہی ںکہ بیض رد تک اد ب موی ہے اورشفق تک زیادتی کی بے 
ہوئی ہاو ری طور پازروا انگ ے1 اہی وت ہو سک وت ڑا لیگ مکادا نون پر 
بھگا۔ ٹر دہ بات جو ہجار ےکلا کی ا مکی ہد ہے جوا سے پ دز ری ےم اکر لی لعل یلم نے ارشاوفر ا 
ٹا میں عصبا تکالیا ظط یتف بی کے ضی رہوگ اح گا کے ار یعصد تک یبد دا ان 
کی ترحیب ہو ہےادردو رکا حص قرب کے مکی وج ےجب ہو جا ۓگا- 











فیوضات رضویه (یلم) ےا٢4‏ 
ولا بیتان اح کے تقدارو ںکایان 
لامور اش یی علیہ ارح ہک ہیں ۔قراب تک وع سے دلایت ععب تفہ کے لیے ہےشنی دومردجم سوا سے 
قرابت کسی عور تک وساطت سے نہ ہو یا وھ وک وو وار ٹکہ ڈوگی الفرشش کے بعد جو ہد تلق 
لفرپش نہہوں 2 ساراءال با نے۔اسیاقرابت دای ہے اور یہا ںبھی دی ترحی و سے جووراظ شت یس مجر ےستتی سب 
میس تم بنا کر ہت گر یرت اہن یشت کا فاص ہوہ یرنہ ہو ں ایاپ پجرداداہ ری دادا وغی رہم اصو لاگ چک یشت اوھ 








وہ تی بھئی ولا بعائی تی بھائی کیا رس تیے بائی کیا ھت چا رسلا اب ری چا کا اھر 
سو تی چیا کاب با پک تی چا سو لا با پھر اپ کےتتقی پا کامنا رو تل ا ایا بھردادا تی با بج سو لا 
چا داد س تی اکا نا رو تیلے ہا کابیاے۔ 
: خلاصہ بک خائدان یش سب سے ذیادد تر بکا رش دا جومردء وووی سے اگر بیاضہ ہونذ جوم بی ےکا سے وی 
ل٢ۓکا‏ ہے و نہ ہوتو یر پوت ےکا ادرحصب کے ول بہونے می ا کا آ آزادہوناشرط سےاگرلام ہےذ ا سکوول یتیل ہل 
صورت ٹیل ول وہہوگا جوأس کے بعدوی ہوکاے۔ ۱ 
نی ا کور کے باپ اود ٹیا دداار ٹا اد ہے باپ اورددائش کرس کور تکا شا نکرنا اہی ںکٹرے. 
ہےکہ با پ ای کے بے (متنی افو اے) کوٹیاحکردہےکاجمکررے۔ 
عصب نہ ہوں نز ماں وی ےی زدادگی نی ء بر یٹ بجر اتی نو اہی ؛ بن یی کردا کی 7 ؛ برا ءء گنت 
بن پھرس وی بن پچ راضیافیٰ اتی بن بیدوفوں ایک در جج کے ہیں ءال کے بین وی ربا کی اولادامی خرجحیب سے پر 
چو بی رما موں :پگ رخالہ بر چازادیین :رای ترحیب سے اک اولاد 
. جب رشع دارم جودشہہوں تو مولی الم والا ۃ مت دہ جس کے پ اھ برا لکا اپ شرف باسلام ہوالادد یدرک یاکرال 
کے بیہا لکادارت ہہوگا دوفو نے ایک دوس رےکادار ہو ہش را لیا ہو( بہارہش راجت 1ک تاب انا ) 
علامہعلا الد بن نکی علی ال رم کھت ؤژں- 
ایلیا کے بعد اشاوالم دی ہے شی ج بک رانک طرف سے اے؟ انوں کےا انار ویاگیاہو 
اوراگ راس کےچتلق بکام :ہو ادرنگا گر دیا اچ سلطانیطرف سے پیدم تی اہول ا نے ال کا کات 
کردیاۃ جائزہوگیا_ 
تقاضحی نے اگرسی نا پائدلرکی سے اپنا نا کرات حا بکفیردلی ےہول“ نی اس صورت می ںای وینئیں .گنی پاشاء 
نے کرای کیا یھی ہے دب کے میا ہواادراگ رای نے ا بالفلڈ یکا ناج اپ باپ مال کے سےگردیاقو یی چائکیں۔ 
٠‏ تظاضی کے بو اض کاب ہے ج بک بایشاداسلام نے اض یکذ یا قیاردیا ہوادرقاشی نے اکر ناب کواجازت :کی 











فیوضات رضویه(كم) ‏ .۔. ۸٣ے‏ ۸ 
نا تماما سور ا لکونابکیاہو۔ کو انا کی مکا نیا کرد ےاگ اسم کے باپ دادانے دی تج کی ہو 
٦ر‏ رے بقم ا لکا لگا حکرد ینا الہ اگر و وق جب کاشتداریاما اکم کرک کراب د+و لیے 

(درثتا کاب الواع) " 
تو ٹیب کی شاد کا اباحت شر قرآن ستتءاحاع 

عا یلا کرام ا لکو جا ئزق اریت ہیں مکنش یعت ں شادئی کے لے ہک یکیاھرک یں کرای مر ےک اک شادود 
گا جاے .ا لکاموت الک کاب اون کرئ مل ال علی بل ہک سضتاودا ٹم کےاجھا یش ہے ۔ 

ا ال ھا نہوتھالیکافرمان ے ) اوتہاری ئورتقں مج سے وو جوٗیس سے اامیہوگئی ہوں ماگ ہیں شب ہو ا نکی 
عدت نین می ہے اور نک بج یجن یں تی ش1 ناشرد ری ضووا ×× )۔(طلان٣)‏ 

یآ تک/ یدال‌ بدا دا ت کر ےجس مس ہم بج کرد ہے ہیںءاورا لآ یت ال طلاق شد و کور تک 
عدت جیان+ہولی ہے جھابھی گی ہواوراے یف ناحی شر نیس ہوا : 

امام وی رای رکچ ہیں :( اودہ وف رتس جنہیں بھی نیش نی سآیا) .یی د وٹ ع رک جنہیں ابی تی یا یفہیں :7 

ا نکی عدتکگھی جن ارہ ۔(تقی راب ؤ۸ت۵۲۷۳۲): . 

اوران تم کچ ہیں ۔ اس گور تک عدت شےجی کی ؟ : ال مور تک د میں ہیں :ایک فو دہ وٹ عم رکی جے بھی 
یٹ آیامیکیس؛اورددسرکی دہ کی ری ارت جو سے اامیدہوگی ے .چا را جاندوتھا ی بے ان درڑوں ریا کورتوں 
کیاعدت میا نکرتے ہوم فمایا اوجہاری‌گورقوں مس سے دو جوئیش سے ا امیر ہوکئی ول ہاگ میں شب ہوا نکی عرت 
ین شپنے ہےءاورا نک بھی جنیں تی ش1 نا رو رائی نہ +واہھ شی ا نکی عدت گیا ای مر ہے۔ 

(زارال ماد هد خرال ماد( 5 / ۔( 595 ) ۔ 

رت عائشر یی او تل عنہایا نر ہی کہ " : یکرگ لعل یلم نے ان سے شاد ںک تا نکی ھرابھی چ ہیں 
تھی اود جب یف ہو گ2 دوف ہر لکیائیس ماوفو ہیس دی دن کریملی ال عفی یلم کے ساتھدہیں۔ 

۱ ( جج ہغاری میٹ( 4940 ) گی لم سیٹبر(.(1499) 

علاء کے قول کے مطابق اس چوٹی ع رآ رکیل یک شادکی ا کا با پک یگ باپ کے علادہوکوئی اورو ینمی سکرسکما اور ال 
ا۶ے سیل یی یت : 

عود تک ا جات کے بخیرکوئ یھی عور کی شادیپی ںکرسکت/ جاک نیکم صلی ا علی یلم لن ےم دیا ہے اوراگر وہ 
اسے ناپپندرکر ےو اسے ثاپجیو نیا ںکرسکت بین پچھوٹی عم رک یکنواری ہگ یکو ہا کی اد ا کا ول دکر کاو دا لکوا از کا 
نیس( جو التاری( 2و روو) ۔ ٠‏ 








فیوضات رضویه (ثمػم) (٥ب4۷‏ 
ا پکیلی عد ا جازت صترہ پر اجما کایان 


علامرای نعبدالبررحم راد دک ہیں * خلا کرام مکا اس پراجھا مہ ےکہ باپ ابق چو پر پچ یکی شادییکریسکتا ہے اوراس 


میں ا سے پگی سےمخودوکر ن ےکی ض ود میس کیو رسو لکرمی لی ارڈ علیہ یلم نے ماشہ بدت اوک شی الڈرتال یما ے شاک 
کی نا نکیع رئیا چھ یاسات بر فیا ءا نایا ان کے والد نے ٹیک می علیہ دیلم ےکیاتھا۔ 
(اگکار(ج 16/ .(49-50) 

اورعلا راہ نج رستقلا لی رص ائش رک ہیں ۔چچوٹی :یکا ادا کی شماد کر پیااس پرانفاقی ہے خلاف شاذقولل کے ۔کیگلہ 
ای باقاق ہے۔(مۃالبارل(۳۳۰۷۶۹۴) ٰ 
بچول یکیرصحیاوداس سے دخو لکر 

عقرناعکرنے سے بی جچزلازعشآل سس سو کسی گار اھکر 
اس سےا لکادخول لا زی تاءاورال لکا ودک دضاحت سے بیان ا ط رم ہوسکنا کہ : 

چض اوقات قاع کے بعد اود وخول مینی جصحی کنل بی طلاق ہو اتی ہے :تاس صورت می انل کے بجھا کا ھی 
ہیں اور بیاپ نموم کے انقبار ےت وٹ عرکی پگ یھی شائل ہے اگ ربمن رکیاگیا نوا سے نص فہراداکرنا ہوگا ادا یک کو 
عد تی ہگ . 

نیف رک ےتیل ال ہمان دتھالیکافر مان ے ۰ اوراگرقم نیس تچھونے سے پیل یا لا دے دواورغم نے ا نکامہریھی 
مقر رکردیا ہے مقر رکگرد٥وم‏ رکا 1آ دھامردے دوہ بیاود بات جےگردوخودسا فکر دی یاو ٹنم جس کے اتھمیش میا حعکیگ رد ے 
وومحافکردے(البقر8( )287 ا درد ورک عورت نیقی بس بعد یں کے تلق ارشھاد با ری تھا ے :) اےامان 
والو جبم من ئورنوں ے نا حکر پھر ات لگانے سے پیل طلاقی دے دوق ان پتہاراكوِلض عد تکا نال ےم شارکروہ 
چا پ۳ دنہ یں درے وواور عیطم یی ےی رفس تکردو( 7اپ( ۔(و4) 

ابس ہنا پر جس توٹی پگ یکا نیا ہو جا تذاسے ناو کے سپ رداس وق تنم کیا جائگا ج بتک دو تی اورمبنشرت کے 
قایلی نی ہو اق ءاوداس ین اس کے پا ون ےکی ش رط نی ؛ جک ہرمیاشر تک بر داش تکر ن ےکی طاقت ہولی اہ اوراگر 
می ہونے کے بلاق وا کی عدت جن ما گی وپ ان ہوا .اس سلہل یی علاء کے یاقوال ہیں جک بل 
گی سےا تا ماس ےو لک اما نرنے وا ل ےکا ردٹیں ۔ 

اما و دی رح ال کے ہیں ! :وٹین کین کی شی ادا سے وخولکاوقت یرک رفا وداورولاسی ای چز 
پک ہوئے ہوں جس می پچوئ بکوقنان:اویض رت اس پگ کیا ایا داداگران م اشتلاف +وقما مات اددا وی کت 








فیوضات رضویه (جلنم) 

تی کہ :فور کی پگ یکواس بیو رکیا ہاگ یکن اس سے جچےوئی بیس . 3 
آورامام شان اور الک اورابوحضیف ہما کے ہیں ۔ ا لکی عد جا برداش تک رن ےکی استطاعت ہے اور یچ زوروں 

م شف ہولی ہے اس ہ کرک تنس گائی مکی درس بھی بجی ہے او رجا کش شی ای عنہا کی حدیٹ . 
خی :اورنہجی اس می عکیاگیا لا ےک کرو دا عمر کنل استطاعت کھتی ہوا کی یی کی جات گی .اورندہی ای 
وت ا سس ےت ےت داودگی راپ کے ہیں عا سیت 
تھایعنہایہت ہت جوان ہوڈتھیں_(شرس سم( و ء.( 206 ) 
صاحب را ۓگور تک دلایت ٹل نراہب ار اع 

. احاف کے جب کورت بی رک ہو جاۓ اورصاحب راتے بن جا قذ ال کے با پکاولا یٹم ہو انی ہے+ اس طرح 


.دہ چا پیندکرے جہاں ا سکوکوئی خوف وخطرد ہوردککی ہےەاورخیورت( مطلق یایدہ) کواپنے اتد اسی صصورت میں رکا 


جاسکا ہے جب امن نہہواورتط ول ہو روالد یا دادااے اپ اتور کےگولیاو ریس ؛ابق راس می یکا سے _ 
اور گی کے ہیں :عورت کے بارے شی نیہ ےکہال لکی پروی اور دک بھال جا رہ ےکی ءشیکہشاد مینتفی 


۰ ولا یت ہوگی اور جنپ خماون کے پا لی جا ےتومردلایتأخ ہوگی- 


اورشا فی کے ہاں بی ےکہ :جب یبال دجاےتذ ا لک ولا یٹم ہوجائی ہے ا ہے دولرکی ہو الڑکا ۔ 
ادرضاللہ کے اں یی ےکہ :اگرلڑکی ہوقددطامد ہیل دوک اوراس کے وال وا ےےعغ رن غکاحن عائسل ہے 1کیونک ای 
حالت یل دش ہ ےکا کے پا کوک ایا ص7 جاۓ جواسے غلط راہ پر لگا اورشر ا بکردے؛اورائ رح ال کی اورال 
کے خاندان پان جائے رگراک ڑا والدہوی کے دارفا ران الوں کے لیے ا ےئ کرنے ای ال سے 
(الموسوعة الفقھیة ( 8 / .( 205 - 204) 
ٍ وس رت سو سی مرو سا یبا پا قاق تی 
ےل کی برا کے گھروالو ںکی ذمہداری جاری رق ہے پا ہے دہ با گی و جائۓ ۷او رھ نے ا لکی شھادکی بہونے پر ذمہ 
دارم ہو ے اکا کیک اذ کے بعد کا اون وم دوجو ود نے ب شر ط لگا گی ج ےک رد ہن دای تہ 
نیا چھاں ا کوک خر ہز جج : 
دلا یت تلاح کے اطلا ق میں فت شا گرتکرن “٠<‏ 
.امام شاف یکا مونف بے ہے ولا یت کاعقی دی کی نیا شغخقت اورم رای ا 6 یر 5" 


ہج لے وك سا اناد ےار ایی : 














7" - 
ت ہناش مگ ۔‫ ۱ ۱ 
نے موق کک تا خی امام شا نل جن کرتے ہیں :می وعہ ہے :باپ اوردادا کے علاد وی دراو نیا وع 
اور ہلغ کی کے مال میں ترفن لک رسکتا۔حالاکمہما لکی حیثیت'ذات کے متا بے مہ کم ہوٹی ہے و بچھرذات کے پا دے 
می تر کر نے کان اپ داد اکےعلاو وی اورک ےد جا سکناے۔ 
۱ ہار دلل سے ہے بنف سی قرابت (ر شی دای ) شفقت اور رق ت کا تقاض اکر گی اس لے اپ ادددادای رح نگ 
' ررشت دارو ںکودلا ی تکاعقن حاصل ہوا اکر ترابتکاپپلدان م بھی سوجود ےن نکیوک ددسرے رش داروں مش اپ اود 
زار ےگ شفقت پا جال ہے۔ا لے جم اپ داد کول یت الا مچھی د پے ہی ]نی ا نک کیا ہواعقدلا زم ہوگا' سے دہ نبا 


لاپ لڑکیبالغ ہونے کے بعد نی ںکر تاس نے مخلاف دمگررشت دارنباغ لک پالڑکیکا نیا مک یلت ہیں لیکن اس 


الو سے پلک کہ بل ہونے پ بیاغیرحامل وگااگر دہ چا یں ذاش نا غکوکزدیں۔ ۱ 

امام شف نے ناب مس پاپ اوردادا کے علاوہ دنر رشتزدارو ںک ا می ولا تکو مال مل ولاعت پا کیا تھا۔ 
مصنف ف ماتے ہیں: مال مل تصر ف کر ن ےکی صصورت اس لف نے کیک اس تصرف می جرد ایا اتا ہے اورتضرف کے 
تج ہیس میں1 نے وا نل ل کر ارکٹمک نیس ہوتا۔ اس لئ اس میس وج ولا یت مفید غاب ت ہیکت ےجس مس الام (لام) 
رن ےکا چب بایا جا تہ تق کیونکہ باپ اورداداکے لاو درد شتے وارو ںکوولا یت الڑا ََ حارکویجتاس لئے ال 
میں ضر ف کا عال اد یکا اکوئی نا اکدویں ہوتا۔ ۰ 


او کا ا :ہکا نے نمز دی ول ت کات دن ےکی وج 


:ان ون ے یسام شی کے نز یک کیاوک اکر ودناہے سان ش انی اپنے مت فک تاحیریش می دحل تل 
کرت ہیں ہتقل اریم ہوا ایک پاففی معالمہ ہے اود جب لی یہ ہو جاے ق ال کے ذر بے ا نل اورجربےکانمبدرج جانا 
ہے مکی ہے : ہم اس نا بالغلڑکی کے یہو نے پگ کی یھ کیہ شی راع مردے قائ ہو چا تاس لے دواچا 
فان خور یکن ادا کے لےمی دو ر ےک دیدرت بای رق سالہذائیہفواہ با لغ انا ہوای 
پہولا یت کات یک یکو حاصل یڑل ہوگاں 

احاف ہی دٹیل پیٹ کر تے ہیں: ولابی کا مدار دو چزوں پر ہوتا ہے۔ضرورت او رکائل شخقت ٢‏ پان کے اور ابا لڑکی 
و یس تھے یلست مھت 
بات خابت ہوگی خواووولکی پا ان اج 

امام شا یکا یکنا رد کےس ات وق توم ہنے ہے جم یدارا اود کے لے ولا تک ضررت 
ا یس رنتی ماس بات لی کرتے تم :ا کی وجر یہ سے :نا با لغ کی می تحبوت سوج یس جنوتی اہو تکی عدممو جو وگ یکی 








بات نے 


فیوضات رضویه (ملثم) 
یب ے مرد کے سا علق ہونا پان ہونا اس کے لج کیا حیثیت رکتا ہے اس لے ب٥نتی‏ الک یک کب بو چس اضانے کا 
باعشڈیس نما ے۔ 
مگاو ہے :ولا یت کے بارے می پاکرہ ہو ےکی ہجاۓ نا با ون ےکا ابا کرت ہیں ۔ ہا مصنف نے بات 
میا نکی ہے :کم نے پاپ دادا کےعلادو درد شتے دارو ںکونا با کیک نیا عکردان کا جو دیا سے ان کی اعد می اکر پیل 
کےا فان کے ذ ری ہوتی ہے کا گحصیات کے یردہوگا' معنف نے یہ بات جیا نکیا ہے :نا اکرمپلگ” نے یہ بات 
ملق طو پرارشاوفمائی ہے اس می سکوئی لیس ہےلش لا ںکو برق ہوگاادرفلا لکوس ہوگا کیو رخص رشن دارخل تم 
کے وت ہیں ق اس کے پارے میں مصنف نے یراول جیا نکیاہے ان یش ولا ی تکاط اتی ترجمیب سے ہوگا جس تجحیب کے 
مطای دوعصہررشۓ داروراشت کےق داار نے ہیں اوروراخ تکیطر, اآثاا می بھی تر بی عصبرددر کے عحص ویو بکرد ےگا 2 
ابا لڑ کے پالیکو با ہ نے کے بعد نے وانےافقیا اگ 
گال ر فإن ررَحَهتَ اب وَالْجَدُم بَعیی الصَفیر وَالصُؤرَۃر قلا یب رَلَهَمَ بن 
ُيهمَا ) ھت کَایلا الرای وَفرَا المَتقََ فَیْلْرَمْ الْعَقّةيمبَاشَرَِهَا كُمَا إذَا بَاشَرَاۂ 
يِرِشَامَاية الو غ ر ون رَرَجَهمَا عَر اب وَالمَة لکل اد بَنهع اترك 
بَلَعء إِنْ شَاءََقَامَعَلَی النگاج و شَاءَكَسَع) رَمَدَاعِنْة بی عَييفَة وَتْحَمَِ 
رَحمَهُمَا الله وَقالَ ابو یُوشٌت رَجمَة الله :کا ِب رَلَهَا اغیتارا بااب وَاأجڈ, : 








وَلَْم اي تَر/0ة اج تَافَصَۃوَالنَفْصَائ بُذوز فور الشَقَقة لتَكرَق العَللِلی 
الْْمَقَاصِد عَتٌی وَالدَارّكُ مُمْنْ بغیار الِذرَاككِء رََِلا الْكَوَابِ فی عَيْر الب 
وَالْکَۂ یتو لم وَالْفَاضضی مُو الصَّوِیخ من الروَاَةلِنسُور اَی فی اَعَيِهمَا 


وَلفْصَان الشَفَقَ فی الاخر قیتخیر . 





رجہ 
پش اگ باپ یاداداان دفول کی شادیکردیے ہیں تاغل کےاود با نل کی ان دوفو کے با ئن ہونے کے بعد 
ان دو ںکوا ےش مرن ےکا افیارش ہوگا کیوئکہ وو دوٹو ںکائل رائۓ رھت میں اورزیادوشغقت رکۓ ہیں نان دیو ںکی 
موجودکی کی وج عق لا زم وجا ۓگا جیا ایا پڑ کےا وی کے باوخت بے بعدرضامند یک بجے یلام +وچاتا_ 
اگرہا پ یاداداکے علا1ہکوگی اور( یش وار )ا نکی شادیکرد تاج نان دول ش سے رای کو( میا ںکوٹ خ مکرن ےکا ۲ 











حوحت۔ جھسو کی چجت شیشجچ ھت تا ١‏ 
فیوضات رضویه (مِلكم) 4۳۶۳ تشریحات عدايه 
رس وقت اخقیارعائل ہوا جبدہ ان بوجائۓ اگر٥ہ‏ اہ میا ںکوبرقرارر ےگا اکر ا ہق ککردے۔ بیراۓ انام 
وو طیفہادداما چجھ کے ند یک ہے سامامالولیسف فرماتے ہیں :ان دوفو ںکوگوگی اق حا ٹیس ہوگا ۔انوں نے اس بھی پاپ 
اوردادا رتا لگیا ہے۔ائن دوفو عفرا ت (س[ امام ابویفادرامام تج کی ویل ہہ ہے : بھائ کی رت داری ئک ہوتی ےاور 
کی شذفقت می کیا ساس دلائی سے جس کے نج می مقاص می قل لکاامکان در ےا زا کان ارک صرف پان ہونے پہ 
ارد ے 5 اکن ہے پیم کےہلقی ہونے میس باپاداداکے علادو ماں اورموض بھی شائل ہوں گے اوری تع رایت 
ے کینکہان یش سے ایک را ۓےکنردرہوتی ہےاوردوسرے می شفق تک کی پالی جا ہے ای تصورت میں الکو خقیاردیا 
جاےگا۔ ۱ 
بلوغ ایاعلاصت ڈغ ہن کامیان 
لڑکے کے با گن ہدن ےکی علاصت کہا ںکواضام ہونے گے اوراس می مور تکوھا کر دی ےکا صلاحیت پیا ھجاۓے 
اوراغزال ہویکت ہو۔ ایل ڑکی کے با ہون ےکی علاصت ہہ ےک ال کو ماہوریی؟ جا اورا شلام ہوجاۓ اورای کے“ ل 
ہوک ہواگر یہ اتیل ن پل ایق پھر جب کے اوولڑکی دوفو ںکا عم رچنددہ سا لکی ہو جا تو وہ ہلغ ےم می دائل ہو 
یں گکی۱ مق بر پلڑکے کے ال ہون ےکک کت ادرک ھرہےادلی کے با ون ےکک ےک مت 
ور‌ے۔ 
را لڑی با ہونے یترب ہوں اوردو ین کہم با ہو نے ہی قذان دنو کی اس بات کت ا ھا جا ےگا اوردھ 
دوفو عم یی با کی مار ہوں گے۔ 
رت اب نگ رکیتے ہی سک یتین ججرکی شی نغزدواحد کے وت پر جہارٹس جانے کے لۓ چھرسو لک ربسلی لعل یلم کے 
سان پیک یاگیاج بک میرک عم چودوسا لج یر حضررت لی ا علیہ ویلم نے بے دای کر دیا نی جہادی رت کے لئے 
یکن نے گے ) پھرخزدہضندق کے موق پہ ج بک ہمیرک عربندوسا لی چھےہ حضررتملی ال علیہ یلم کے سا رن پیک یاگیاتھ ۱ 
پی٥لی‏ ان علیہ قلم نے چجھے جہادیٹش جان ےکی اجازت عطاءف ماد کیوکنہ با ون ےک عم رچندروسال سے ) فرتعم رین 
عہدالزیفرماتے ہی ںکیگرلڑ نے والوں اوراڑکوں کے درمیان خر قکر نیدالی ے(ہفاریسل کک وش ریف رح ۳ءحد یٹ ؛۷٥۵)‏ 
جب ححفتعمرہ ن عبدال زین نے یبحدی کات ذکودہ با ج”ملرارشادف با اکس سےا نک مرادین یک جب لڑکاپچددہ - 
س بت سی چکعئئی کم 
پلرمال ے- 











فیوضات رضویه (جلشم) 
ما یی ایور کانتی لم 

ان لڑکی یالڑ کےکابوفت س ےل ولی کے کی ہوئے ہیا عکو ال ہونے پردوکر دی ےکا اخقیار ضیار بل کہلاتا ہے۔ 
اسلام نے خوا ٥‏ نکوابزدوای تقوقی عطاکرتے ہوئۓ خیار بد کات عطا کیا جھاسلام کے نز یک انقرادگی تقذقی کے باب ٹس 
زی احقیارکی حقیت رکنتاہے۔احاف کے زد یک اگ ری ولینے با باغ کے پالڑک یکا کیا ہقد ہا یلاگ ان ہونے پر 

۱ خیا ریغ ای استوا لیک کے کا عش مک بت ہیں۔ 

شع با خاقو نکوریاحقیار ال ہک کروی نے ا سکیا جاز ت کے دفی را کا کا کیا ہو حدم رض اک نا پاے 
اس کا ئکوشلیم نک نے اود ہا اق ارد ےکا خقیار حاصصل ہےء ای طر ایک نال ےکویھی٘ش کا نا انی کے ز مانہرش کسی دی 
ن ےکیا ہو یلو ا کے بعدعدم رضا کی بنا ء پر شیا بورغ حاکل ے- . 

خیار ہاو کےت نکی مناءپرمعفرتحبدانشر بن گ رش ابر سے مردئیا ایک عد بیت مبادکہ ےجنس می راہن مظعون 
نے ای یی اورحرت ئشان من عو نکی صاحب زار کا اح خلت اللہ ن ررش اللہ عنمماےکرد پا تھا اوروولڑکی 
یوقت نیا ن انی . بوفت کے بعد سلڑکی نے تضوربی ٠‏ سای لی کی خدست یش عاضوکرای جوا ع کلم 
کرنے ےا گا رکردیا۔ ۱ 

. ضر تئپرایٹد بک گر نال ماے رد رشان بیو نات ہوئےاور ہما نگان شوہ مین 
امیہبن عارش بن ا سے ایک بی جچھوڈڑی اورالیے بھائی را من مظ انکووی کی ۔ راوگ عبدانشہ سک ؤں :یپدیڈں 
میرے خالو جھے۔ میں نے راہ ین ظعو نکوغثان بن مو نکی بٹی سے مکاح کا پیا مکشہجا 2ال نے میرافکا ال سےگرادیا 
اس کے بعد خرن شع ہا ڑی ای مال کے پا آبااوراے مال کال دیا۔ددگورت ا کی شرف مال ہو اوک یی اپ 
ایک رف اپ :گر دس نے ار انا کا سال راغلی دا لمکا 
یس شی ہواں۔ 

رام من عون نے عت کیا :یارسول اللہ ابریرے بھائ یک : اور رے بھائینے بے اس ک ےنتا بعی تک 
یٹس مم ا کی شادیی اس کے ما موں ذادکبد ان بن گر ےکردی۔ می نے ا لک ھلاگی اورکغو می کوٹ یھی نہکی لیکن ہے 
عورت اپقی ما کی خوائپ کی طرف مال ہوئی اس پررسول ار صلی اش علیہ دآلہ دی نے فرمایا :دہشم ہےلنداا کا مکاح اس 
گی اجازت کے بفیڑکو سکیا جاسکتا راو یکتے ہیں زاس کے یراس کے الکن ےکا جنگڑاہ ینم ہوگیاادرا نے مفیرہ سے 
شادیکرکی۔(اھر ینیل :سور بت٣۷‏ ۱۷۳) 

یس حضوربی 1کری مس اف عل :لہ لم نے ا کی اح یکا دیالودفر مایا :سی یو کا نان کےا از ٹن کے ا کیا 
جاتے بی اگردوخاموش ہیں ند دی ا نکی اازت ہے۔( پت باسضنکبری.1241 : 7) : 

۰ :_ ہے و 











فیوضات رضویه (جلٹم) تشریحات هدايه 





حضرتئبدا بن ما سے ددایت ہ ےک رای ککنواریالکی نکی غرمت یں حا ہوتی اور وٹ یکا کے 
کی می کے ایا کا نا کر دا ہے تن یملی الف علیہ دآلہ یلم نے ا سکواخقیار دا(لشنی آمردہ اہن نع تعکر 
رے)۔( تمعن ابد دا ود: جلددوم :عد یتگر 01" 
زخوئی بلوخغت میں ول مدگیقجو لکیاجا ۓگا 
۱ علام عل الین مکی علیرا کرحم کے می ںک راگ یڑک یکا نیا ا بائ ہوک راس کے پاپ نےکر دیاد ہی ہے می پالغہہول 
میرا ا نچ نہہواادرا ںکاباپ اش رہن ہے نبال ہے ادر ٹاک ہےتذ اکر لکیامرف بر لکی ہوادرمربقہ (8 بر لع رتقریبا 
“)ولک یکاقول انا جا ۓگااوداگر دوفو نے اپنے اپنے وو ے پرگواوڈیٹی سیے تو لغ کےگوا تر بی ہے ۔ ناکرا کے مراتقی 
(۲ سا لتق یاعرہو )نے اپ بورغ کا وو کیا تا یکاقول متجرمے :فلا اس کے باپ نے اک یکوئی ےڈا :یہن ہے 
میں پا ہوں اورگ 00 ا ںکا اپ ماخ یدارکہتا ہے :ابا لغ ہےت با لغ ہوناقرار پا ےاج ب کہا کی عمرا فا ہو۔ 
(درختارءکتاب النکاع :ن٣‏ جل۵٦۱ء‏ بیردت ) 
.مج جیا کے افقضیار یس اض کے تین کی ش رطذکابیان 
٠‏ وَمْ رتمک اعت َلهّذ یَنْمَل الگ وَالڈنّی مل لزان فی ث الاحَرِ قبِفْکَرالی 
سام .وَعتَاز الْودي لتفع مَرَر عَلِیْوَهورَِكة ال لها ر وَإِكَذ يَعْتَسُ 
بالنتی َاغْْر تَا وَالاَفما َقَتقْر لی الْقَسَاع) 
رج 
ات دوراس پارے یش تاضیکافیصلشریاقراردیگیاہے یذ اوکرنے کے انی اعم اس کے بخلاف ہے یندا پہ 
2 رن ضر رکودورکرنے کے لئے جوضررٹفی ےاو ربخ لاکن ہونا ہے۔ ای لیے ہاو رمث دوفو ںکوشائل ہوگاں نیل 
اے دو میٹ ککوتق یں الزا قراردیا جا ےگا ای کےتی تاج ہوگا۔ جہا ں ک7 زاوکر نے کےانقیا را ے 
تو ودوائع ض رکودورکرنے کے لج ہاورووا: کورت مکی تکاز یادہ ہونا ہے مچی وجہ ہے :اسے انان سے۔اتینت سکیاگیا 
اذ اس انقبارسے دورکر مج رہوگااوردورکرنے میں ای کے تیلےکی اض ور تی ہوڈی۔ 
شر : ٠‏ 
صاحب پرایرنے بیمتلہبیا نکیاے: جس نا پالغٹ کے الیکا حا باپ یا داداکعلا وی اوٹ شی مز نکیا ہواے 
ان ہونے سے بدا عکوڑ کر کا ا تیر ح۔اصل ہوا ہےاس کے لئ اض یکافیصل بضروری سے کیون ازخودتماصضی کےمیچملے کے 


٦ چ‎ _  ےے۔ےس‎ 








[ فیرضات رضویه (بلٹ) (4۳۷ 
پخی راغ قرائکیں دباجالکتا۔ 

ای پر رات اف لکیا اتا :اگ رکوکی عور تکیی ہو سی گرا ےآ زاکردیاجائے فو اس ےگھگ اپ لا کون 
کر نے کااختیا ہوا ہے اوراس انار کے لئے قاضی کے نیل ہی ضرور یٹنیس ہو ؟ 

مصنف نے ا لکاجواب بیدا :یہاں شی نا بالغ لی پالڑ کے کے با ہونے پر لے وا لے افقیاریس پیشید ڑل لکورور 
کرنا ہے اورحی وج ہے :اتا ذرکراوسونف دوفو لکوحاصل ہوتا ہے نس صورت بل دوصرے یس سیت می الام فرارریا 
جا ےگا سجن ” بس دن نا با لغ ہونے کے عالم یں ا کا میا حعکیاخھاال نے مناسب رش کا یل کیل رکھا تال بارے بل 
اش کے یل ہک ضردرت ہوگی جآ زادہونے پرکنیکو لے ول اختاراس ن لف ے یوک ددایک ایل ذو رکرنے کے 
لئے ہے جودام اورفضایاں ہے ادددہ ہی ہے :نٹ ہرک کورت پرکلیت زیادہ ہو جا ۓےگ لن پل دو دوطلاقو کا مالک ک تھا اب دو تین 
لو کاب تک ہوچا ۓگا_ 

کی وجہ ہے :آ زادہونے پر لیے والا یا ختارگورت کے ساتیخصوش ماس لے اس میں شوہرکو لے دالے اضائی ایارک 
پ ےکر نے کا مم پایاجا ےگا اورا پیا ذات ےک انقصا نکودورکرنۓے کے لئے اض کے یلک ضردرتکیں ہوئی ا 
نپا لی کےاخیار ناک مدرتکامیان 

نت رن لنٹ اشَیرَا لاق پگ کٹ لَرَم و و ارک 

لاح ة قَلي اھر تی و ہت 4 شَرَط الْيلم بأصْلِ گاج تا تنگ 

يِنٰ السضَوّفِ ال رد ء َالوَلی رڈ یه قَغفِرَث بالْجَهُلِ ء ء وم بُفَرَط الم بِالِبار 

حََرغ من لو اکم رع ول دز ایل لِم ؛ پولانی 

لقن ٥لا‏ تفَرغ ِممِلیَالَعدر بالمَهُلِ وت اجار ۔ 
تر جم ٠‏ 
0 کے بحعدصاتین کے دیک جب دنا با کی با ہو جا اوراے اکا کاعلم ہواوروہ امس ر ہے فو را لگا 
رضا من دشار ہوگی' لیکن اگر اے نیاح اعم نہ بچھراے اس وق ت کک افقیارحاصل ہوگاج بکک اس مکی چا اوروہ 
خا یکس درلقی مم دن ےکی شر ط ال نیا کے بارے یش ہے کیوکردوتضرف رف ائی کے بارے می سکرستی ہے(اوراییا 
ہکا ہے ) اکر اس بارے ہیل می ا سکاؤیا ںکرنے کے پارے یس مقر ہوا درا سک یکم نہ ہو کا ہو قلعم ہونے 
گی و سے مع درشار موی ۔ یہاں پر انقیار ہے“ “اعم ہو غکوش ماق نی دیایاکیونکہودلکی ا ا نشی اکا مکی 
مخت حا لکرحکی بی دواسلائی ریاست میں روری ہت لام ہون ےکی وجہ سے اسے موقر ایل دیا چاستا اس کے 


: اہ 





ا[ فیں ضات رضویه (لاكم) 
برخلا فآ زادہونے وا کیٹ امم ہے ا ا ا 
یہ سےاے مڈورقرا رقراردیاجاساے- 
علامیی بک نگ بیدگ تی لیر کت یں۔ 
عور کور متلوم نر اکراسے خیار بد حاصل ہے اس بناب ئل نے اس یلد رآ بھی کیا اب اسے بی متلمعلوم ہوا 
۱ اب پیو سک رک یراس کے لی تل خی اوداون کسی کے خیاح یش ہے ابآ زادہوئی ت2 اسے خیا رق حاصل ےک بعد 
آ زادیی اہ ا ماپ بای رےیا کے ال کے یجول عذر ےک انیو کوک سیکا موڈنہس اوھ وہر 
ا وت عاضصل اون یھنا خودایکاتصورےلپڑا قائل مجزوریٹل یل رکا یا غیب پالغ ہو ےق لوت سے خیاریلوغ اط نہ+وگا 
ج بتک صاف ود پہاپٹی رضا کوٹ ایافنل جورضاپ ولا تکرےل(مشلا وس لہا کنا ؛م ےناد ینا وی پرداشی ھنم نہ بایا 
جاۓ نیس سے اشھ جانا بھی یرک یی کر کر لکاتتخ رد لکرگر لکادنت .ایال فائ۔ ۔برلانم 
کر ےگا نمی اگمراس سے ڑٹی ضویف میجینیس موم و و ازم ہوگااگر چفرقت 
جابزوجے×۔(جھ ور رہ+“ کاب الیکاع) 
علامہجلا کال بن کی علیہ ال رح کھت ؤں- 
اواگرلی نےےورت با کایائع اس کےسابنےکردیاور ےا کال ھی جوااو کو تکیا تیر ضاے۔ با ام جو گید 
ہرۓ وٹ اقرب کے ہیںءاگر وی بی یائٹی نے وکا کا ادن طل کیا وت انی بل ہاگ ور تک ری ےہ راس 
ان کے الا ظط سی پکوئی ایا لکرے جوقول کےعم می ہور خلا میا فطل بکرنا :خی سے ہس لوت پرراشی ہونا ەمہریا 
فقو لکرن اوراگرولی نے عورت س ےکھاہش بی چاہتاہو ںکیفلاں نے راثیا حکردوں۔ای ان کہا نیک سے جب چلاگ یھ 
٦‏ گی مس اض یں اورد یکا کاملم نہ ہوااد راب کردیاق کچ ہوگیا۔(درتار تاب الگا ع) 
لڑکی اورٹڑ کے کے اخققیار کے اغخام یں ف رق بے ٠‏ 
لع از کر کل کت ء ول ار الام ما پک ریت از تجی؛ 
من تا ْمْلم ا رِص ء وَكَذلِك الْعَا رفا مَعَلبِھَا الزَرْجقبْلَ اناج اعَْیيارا 
دو کازو ا ئیکو الیگاج, وجز للا فیْ عق لِکرلاَنڈ لی انجر 
انعَغلس انت الام ین عق اب لاہ تم کت یت وَج نزک ٰ 


یکا رج 


الْعَليِ فطل رص غَيْرَاََ سُکُوْت الیگر رِضّاء یخلافِ خیَارِ لتق لن لت 


ات المَرْلی رَُر لتاق قَْتبَر فنہ الْمخِلِسُ تَمَاهِیْ حجار الْمَحَیِرَةَء 


ججسے_>__ْ. مم 








فیوضات رضویه (لشم) تشریحات عدايه 





ا 
اور اک ول یکا اخقیارا کی خمامٹی ےم ہو چا ےگا ہبلغ لڑ کےکاا یراس وق تک کشخ نکنس ہوگا جب کک ور 

گنی د اکر داش ہو ںیا کی طرف ےکوئی اڑی چڑسا ے1 جس سے یہ یتہج جا ۓےکمددراشھی ہے۔ای طرع 
دشار تک جب ا لکش ہرال کے با ہونے سے چپ اس کس اج دخو لکر لے۔ا علم کا کےآ ا کی ہلت پر 
تا کیا جا ےگ۔ با ہونے پر عاصل ہدنے وال اخقیار اکر و یقن م رپفل کےا خرکک رقرائشش رہےگ راودا کے ستن 
یرپ اٹھ ان ےکی دجے پا یں ہوگا۔ا لک وجہ یہ ہے: مز وج تکوغاب تکر نے کے لے خا رت نیس ہوا پگ ا لل سے 
مکی وب سے ہے( کی اس کے اتھزیادقی کیک ہوک بی رضامندیی کےساتدجی پا ہوا ہم اکر وک خاسوتی ا سکی 
رضا مندی موی۔1 زادہونے بے حاصل ہونے والا اخقیارانس کے برخلاف ہوگا کیوکہ دہ مولی (آ تام کے اشبات کے ذریے 
ات بواہے اورد ہآ زاوکرنا تاس بارے می یف لکا ایا رکا ا ےگا جم کہا کورت کے بارے ٹس ہوتا ہے یج اتا 
دیاگیاہو۔ 
پاکرو کے تو طاخقار کےفقبی مال 

علام ران عابد بن شی فی عل ار کھت ہیں اورک ول ا کورت سے ودنا کا کر نا چا تا ہے اوراجازت لی ےگیاال 
نے کو تکیا فی دضا ہے اود اگ فیا اپنے س ےکرلیا ا ب ند اورسکو کیا ردد ہے رضا نیس ۔اوراگسی ام کی فہرتے 
عورت تے ان ما گال نے الکارگردیانگردٹی نے ا سے کا ںکردیا۔ اب نج رکٹ اور اکھت دحی تذ ان ہوگیا اوراگ رکا 
ما پیل ھی سےأس ے کا نیل چا ہقی ہو تی رد ہے او راکرس وق تی ھا رکیا بح دکدرضا خاہركة ا جائزن 
ہوا۔ 

اوران لی یل بھی ضروری ہےکررینس سے نیا عکر ن ےکا اداد دا کا نام ال رع لیا جائے جم سکود وکورت جال 
گے۔ ابو ںکہاک ایک مردے تراما کردوں یلو ںک فلا تام سےایگخسش سے نکا کک دو لن پوں اؤ نکش ہوگتا_ اور 
اگ یو ںکہاکفطاں بافطاں سے تی ایا حکردوں اودکورت نے مو کیا تق ان ہوگیا۔ان دوول میں جس ایک سے چا ےکر 
دے بالو ںکہاکہ پا فیس الین میں ےی سے کا حکردوں یایا ںکہاکہ پچازاد بھا ول مل کسی سے اکا حعکردوں اورسکو گیا 
اوران دوڈوں صسورتوں بی ان س بکوجائقیکھی ہونو ان ہوگیا۔سان یس جس ایک س ےک ہکا ہو جا ےگا اورسبکوجانقی نہ ہوقذ ان 
ہیں۔ 

اوراگرثورت نے اپ عام دے دیا ہلا وی غےکہاکہ بہت سے لکول نے پا کہا ہے :کورت کہا جو کرے ہے 
متضکورہے پاٹ ےق چا نا حکرد ےاذ یاان عام ہے جس سے چا ہنا حکرد ےگ را صورت می ںبھی اگرکسی نا نٹ 


و 00ن 








فیوضات رضویه (لاتم) 
کیضبدتعورت یٹترالفارکرچگیا یذ ای کے باارے می ان ند ھا جا گا کرٹ 
ما نے شرط ایا پذااکر ہو جانا ا ےک اختلاف سے پناے اوراگر ذکرزہکیانة رود ےک جوطبرہا باندھاجاے ودمرشل ےکم 
نز ہواورکم ہوا رگورت کےراشی ہو عق تہہوگا۔اوراگرزیاد وی ہول گر چکورت رای ہواوااکواخت ائ کات حائل ہے 
نی ج بک کی یر نے میا کیا ہواورولی نے خوداہ کیا تذابکون :ا عترا کرے ۔(رفتار ع۳ ل1۵۹ جروت ) 
خرار لو سےفرتت کے طلاقی نون کابیان 
و لم مر بَا لزغ لیت بطادو وه يَخُ بن انی ول طلاق لها ء رکذ 


ےن ال مُوَالَِّی مَلکھَا وَهو مَِكَ ٠‏ 





و پھر ہلغ ہونے پرعاصل ہونے والےانقیارکی وہ سے ہونے وا یمرگ طلاقی شا ریس ہگ" کیوکہبیماحدکی خالو نگ 
طرف ےکھی درست ہوتی ےکور تکوطلا قکااخنیازیٹس ہے ۔(کنی رکے پ7 زاوہونے بر حاصل ہونے وائے اتی رکابھی 
یم ےج سک جہنم ما نکر پگ ہیں لیکن جسعور تکوودگ یکا اخنیارد گیا ہا کا معابل ہراس کے برخلاف جے کین ال 
صورت می شوہری نے ا کو ما الک بنایاسے اورشو ری طلاقیکا(اصل پابھی ما کک ہے 

شر 

علا مان ھا بجع شا بی تی علی ارحص ھت ہیں۔ 

اگوی ہوچھی ےت سے بعدکورت کے لے ع بھی ہے درینئیس اورال ز مان وت یں اکرش ہراس طلاقی د ےت ۱ 
اع زیڈوگی اور ین ا فیس با اگ پچ ریس ددنو کاب ہما ہو شو ہین طلا کا باتک ہوگا۔ 

اوراگ ریپ کا مکاح ہواال کے بعد ش ہر کے بیہای سے ہآ ا اس نے لے لیا رض خابت شہہوگی۔ وی اراس کے 
یہا ھا اک کن پا کی خدس تک اور پپلبھی خدمتکرک یت رضائیس .ا بالن خلا کا ا الو ے ان کول ے 
کرد با را نکو زاوکردیا۔ اب بارخ ہو ےنا نکوخیا بد م!صلینیش اوراگرلو یکو زائوکر نے کے بعدر نا کات بالفہ ہو نے 
کے بعداے خیارعاص٥ل‏ ہے۔ (ر تار ءکتاب اکا 
انار اخیارطلا ا یں ہے 

جہاں سے حتف سس ایا رواعتما لکرنے کے مال ڈکرکررہے ہیی ۔انہوں نے ہہ بات جیا نکیا ہے :ہا ہونے ےہ 
لے ولالن کا ایا رطلاق شازکیس ہوگا .رف نے ا سک کی دی ہیما نکیا ے: :بے عور تکیطرف ےبھی ہوسکنا ہے ای 





سے۔۔۔_ مم 











فیوضات رضویه (جلام) ٠‏ 
وے ےہ رہ لیکن 
.کسی عور تک کہا جائۓ ما چا ہی زا تکواخقیا کی ہذاودودارٹی ذاتکواخت کے یہ بات طلاقیشار وو ے_ 
ال لک وجرسہ ہے :ال رع شوہرنے اکور تکواس چڑکایا ٹک مایا ےک رووا ذاتطلاقی د ےکن ہے عالک تفیقت ش 


پرقی طلا کاما لک ےجب دوطلا تی کا لک ن وو سی دوس ر ےکی ا سکاما لک بنا کنا ہے۔ 
جب ابا میا بیدکی یش ےکوی ایک فوت ہوجاۓ 
فئاِن مَات اَعثمتا بل لزغ رَرِك ارہ وَکذا اعت وہ الاو و 
لن آصل انْعَفْد صَِيْح وَالیلْك تب یم وَقڈ الھی بالْمرْتِ, بت 


طول ِا مات اذ ال بل اإجَازۃ کی الیگاع ككَة رت فیطل بلب 











اک ران ددفوں میاں وگ می ےکول لک با ہونے سے پیم رج اق درا ںکادارٹ +دگا ۔۔ ای ط رب اگردہ 

ان نے کے بع دی سے پفوت بوجاحاہےت بھی مب ینک مہوگا سا لیا وہہ ہے :ال کے اعقبارے میق ہے اودال 
کے ذر لیت طابت ہے جومو تک وج سے انام پر ہوئی لگن اکر وی نے اس مال یح لیا و( اس 
نے شاد یکردادیی ہو )ت2 جب رین مس کوک ایک نیا عکو چا زقراردینے سے پ یف ت ہوجا ےل( جک رختلف ہوگا)۔ اس 
کاپجیے: سد مر اگ قرف ہناد ہد کے ہوا یہاں یا واا کر 
ہے منربل پقنہوگیاں 

شب 

یعاد شا یع الک ہں ۔اوداگمر وٹ نے تاج آردیا گور کیٹ کی ای نے سکو کیانگراس وت 
ش ہریر چکاتھا انیل اوراگ رش ہرکے مرجانے کے بھ تی ہ ےکمیرنے اذلنا سے میرے پاپ نے اس سے اکا کیا اور 
شوہ رکے ورشا کا رک بی تو عور تکاقول متا ہاۓےگابزادارٹ ہوک اورعۃ ت داب - او را رگورت نے یپا نگیاک مر رے 
ان کےافی ریا ہواگر جب کا کیٹ کی مر نے نیا حکویا وکیا اب درکاقول مجر اب ضہہ را ےگ نیرٹ ۔دپا 
یکذ تگز ار ےک مان اگر وا می بی بقاعت تگزارے ون لگراک کنا چا توق تکگ ردکی جا گ کہ 
جب اکرانے ابا نیا ہونابیا نکیاقذاب خی وڈ ت کیو رمیا حر ےکی ۔(ر تار تاب النکا ن٣‏ یش ۵ ےاءبیروت ) 











ملا 
ومن لغ لڑر کےا ور پاش کوولا بیت( تصرف )کات یکیں ہوا 
َال رام يد وَلاصََیر زَلمَجُْزن4 لہ لا وِلَانَة لم علی الفْيهمٰ قازلی ان 
۱ تلبُک لی عَيْرِهمْ ون هلذہ وِلَايَةتكرِبَة نکر فی التقویض اِلی موْلاءِ 
ٰ ڑرمہ 
مصضفراتے ہیں فلام نبا لڑ کے نو نکوکوئی ولایت حاصل یں ہوگی ۔اہ کی وع ہہ ہے :ا نلوگ ںکواٹی ذات 
شتآ کے ہرے مں تقر فکرنےناافقیارحاصل نیس ہوتا. می بات زیادہ فی ہ ےک دورد کے بارے م٠‏ بی می بات مات نہ 
ِ ہو۔ ا کی بیوبگی ے:تحر فکا ىیقق شفقت پپڑنی ہے اوران لوگو ںکو یق تفوئی لکرنے می نظ( شخقت )کا لن پیا 
اون 8 ۱ 
شر 
وا یت ال لکول گی جولوگوں می ا کا سب سے ترجا ہےء چا ہے دہ ماں بی وین شر ایر ےک وپٹحکندوہوشیا رہ یہ 
اس بچھوے ےکی دہ بھال تقصود ہے:اورجتون و پانگل اورکن رذ ہ نکی دکیہ بھال ری ہےءلہطہ اجب اس کے رج رشنترداروں 
سکوئی ا سکی دک بھا لکرنے والا ہن دوددسرول سے زیاددمقرارے ۔ ۱ ۱ 
نوا بی تآزاوک رن والو ںکاے 
حقرت ابع رکتے ہی ںکرصو لکریمملی ال علیہ یلم نے فیا بین کسی( مشترک ) غلام کے اپ حصکوآزاد 
کے( تو ہس کے لے پپتر یی جےکہ) اگ راس کے پاس اتا مال موجود ہوجو( اس لام کے باقی تحسون ) یقت کے اق ربھ 
ناف کے ساتھ( یی بفی ری شیٹی کے )اس لام کے( باتی ان تصوں ) کی مت ائی جا گی اور دہ ال غمام کے 
دوسر ےش ریو ںکوان کےتصو کی قیت دے دے ووغلام ا کی طرف سےآ زاد ہو جات ۓےگاو رگ را کے پاس اتا مال شدووقھ 
راس خلا مک جوحص ا ہش نےآ زادکیاےد ہآ زادہد جا ۓےگا( اوردوس رےیشرکاء کے ت ےملک رہیں ے۔ 
( جزاری سک کو زشریں:جلروم:حدیٹہم 574) 
اس حد یکا ا ہرکی لوم اس بات پر ولا تکرا ہ ےک اگ رابک غلام کش دو مالک مہوں اوران یل سےآیک حصردار 
انا ص1 زادکرنا از اگروہآ زاوکرنے وااتف صاحب مقدو ہو وو دص ۔ ےش ری ککوااس کےحصہ کے قد رقیمت اداکردے 
ال صورت مل وو غلاما ا کی طرف ےآ زادہو جا ۓگا اوراگ۲ رآ زاوکرے واانشی صاحب مقدورتہو( اورووص مث ر ریک لا 
اس کے حص یقت اداشدک کیا ہو) تس صورت بی ووظلا ما ہل کے حصہ کے پبقد رنآ زادہو جا ےگا اور دوس ےش رک 
کے ص کے ہبقر خلا ہر ےگا۔ 








ججسے۔۔_۔۔۔.ٍٍ 








فیوضات رضویه (مم) 

نیز حعدی ٹکا ا ہرک لوم اس بات پرد لا تکرتا ےکآ زای اوطلائ یج کی نکی ہیں( می یی خلا کا بھ تصآ زادہو 

جاناادر پوت فلامر ہنا جائزر چا ہے ) اورددس رےیش ری ککوانا جآ زاوکر نے موی سکیا امک ار ضہ اس لام سے اسقرھا 

(محنت) کال جاے انا ےرت ام شال کائی سک بے- 

حضرتاا مم ابوطیفہ با جود یآ زا اودفلائی ککیجزیی ہونےکاقال ہین ال صورت یں ان کا سک بی ے 
اگ رآ زا رکرنے دا صاحب مقدود ہو وود دم ےش ری کات گھردے( مجحی ود ا سکواس کے حص کی آجتاداررے) 
ادوس راشریک اپنے جھے کے بقرراس لام سے استسھا ءکرائے یادہ ش بی کچھی اپنا ہآ زادکرد ہے اود اگ رآ زا وگر نے والانل 
صاحب مقدددتہ+ون روہ اپ ش ری ککوا کا حص بھی ردے۔ نہد ہش کیک یا قذ ا فلام سے استسعاء کے ذر لج راپنے ےکی 
بت ضر لر نے پااپنا صآ زا کرد ےا صورت ین ول دوفو ںکوحاصل ہدگا پا بارےصاتین لشنی حفرت امام الو 
سفاوراما مرکا یل س ےک1 زا وکرنے واااس اک رصاحب مقدور و ہوم ےر ش ری ککاحصہپیردےاوراگرصاحب مقرور 
ہو دوس اش ریک اس فلام سے استستاء کے ذ لیران حص کی قمت عاص٥‏ لک نے ء اور چون ہآ زادیی تج ز نیس ہوثی اس لئے اس 
صصورت یی لف ولا رفآ اوک نے وا ن کو حاصسل ہوگا_ 

صاخجین کےہ فک رٹل یعدمڈے۔ 

او حجٹرت ابو ہیر" نیک رم مملی اش علیہ دم ٹف لک ت ہی ںکآ پل ا علی لم نےفرایا ٹس( ٹیں) 
خلام کے اہ حص کو اکر ےگا دو ظلام پودا آ زادہو جا ۓگ( ایآ ادگ ا لآ زاوگرنے وا ےن کی طرف ےتور 
ہوگی) اوراکرا اٹ کے پل( انھا) مال ہو( کرد واپے حص کے علادہباقی سو ںکی عق تک ادا کہ کات دوسرے 
شرکا ہکان کےتصو ںکی قمت دنے دے ) اوداگراس کے پا انقامال نہ ہوق رہ وخلام( لن اتی تصول ) کے بق رحنت 
مردوگ یاددسرےشرکا وکی خدت پر مامورکیا جائے لیکن فلامکو( کی ال ےکاماو رن تکی ) مشقت می جنلا زکیا چاے( جو 
ا لک طاقت ےپاہرو) - '( بفاری لم کگروخریں جلرسم:حدیٹ ہر 575) 

لاظام لین تہا راف یق لکر تے ہو ےکھت ہیں 

ادرولاگر اگل وکیا تا کی ولایت جاتی دی اوراگ را مکپاکل ہ ےک گی اکر بت ہے او ری شی میلو ولا یت 
اتی ہے+افا ہک حاات می ج پھھ نا تک پیا ناف ہوں گے۔ (عال مگ یرک تاب الا ) 
ولایت کے انال یں اہب ارہ 

راہب ار دہ کیٹھا ءال پیعفخق ہیں اوران می لکوئی اختلافجی سک والمدادرداد ای وفات کے بعد بڑ ھا بہتو کاو لی ہو 
گان وٹ کی تیب مس اا ن کا ختلاف پایا جا ا ہے اس میں اختلا فی سک اگ رلڑ یکاباپ یا دادایا ا یادالدکی انب ے بھی تٰ 
رپس نہو وق ا سکاب ڑابھائی یلک یکا ہوگا۔ 








فیرضات رضویه (طلاٹم) تث ذریحاد مدیں] 

لڑکیکی ولا یت می لک کی شا یکر شا ہےا دای ےی ےی م1 زی سد ک 
نے سک ا جات کےےاخرشاد کن چا ئل :ہی اکب یاں ×پڑاے- 

دوسا ام مانادلای تکاس فابم ےک بے و وٹ 0 
نے ؛اورقام مال معا لات تےکر ناشائل ہیں ءاودیچھو نے ہے اور گی اور جو مال میں تصرف کا یں اس کےس اتنس 
یس ملا ٹن اورکند کن اوداگ رن باھائی ملف ہون ےکی رکا ہو جائے اورٹکی مال م ضس ترف ربھتی وق ا کا مالک 
کےسپ کرد یا جا گا کین راربا تہوتل یکافر مان ے ا 

اورقیو ںکو کو کرد وجب ایا کی رکا جا یں اورق ان میس ہوشیاری اوزنسن تر ہب دیو یں ان کے مال اپ 
دوہ اوران کے پڑے جا نے کے ڈر سے اان کے مال جلری جلدری فضول خرجچیوں میں موم تک۷روہ مال دارو ںکو چا ہے“( ان 
کے مال سے ) یچتےد ہیں ءہاں ملین شتاع ہ وق سور کے مطاق دای طور ےکھا نے :ھجب یں ان کے مالی سو یگوہ نا 
لو دداصل صاب نے وا اڈ تھالی ہی کان ے۔(ضاء۵۷) 

پبھائی کے لییے ہکن کے مال بیس سے اہ کی رضامندی کے فی بھی یہنا ج یں سے .ان اموال اوس پروی اوریگران 
نے ایس می کل و بلوعف تک ش رط ہوا ضرورک ہے اس ےکی چئ اورجنون کے دک ی تی ہگ لشنی دہ وی یں بن 
میں 

میہاں جحیی کے لیے ای کگز اش سے :سی ولا یت باپ سے داداکی طرف دو پھر بائ کی ط رف یئل ہولی ہے “نین 
می ولا یت شس اولا کی ترحیب یس اختلا فکاکوڈتحلن٠یسں-‏ 

ااف کے ہاں اپ اد رای نے جس کی وص تکی ہواد رر داد و راس نے کی شس تگ ہدارا اورائی 
نے کی وی تک بوومی ہوگا۔ 

مکی أدرخایل کے ہاں باپ اور پھر لکی جانب سے وع تکرد ہن او رای با یکا قائم امس دی ۓگ ۔ 

اورشانی نطرات کے ہاں باپ اورپگرداداچران مس اق ر تن وان ےکی جانب سے جع تکرد ٹس برای با کا ۶م 
امن ول ےگا 

عقاقٍل :ال ولا یت اپ ادردادا کے بعد مال کے لیے ہوگی اویچ اس کے بعداترب تر بن حص نس کے رات ا امام اتد 
ے ایک رداتإدے۔(الا٘صاف( 75( 324) 
اذہ سکوسلمان پروابیت عاصل یش ول 

طر4 وِلَاَة لانگافر علی لہ لِقَرْاے تَعَاٰی <وَكَنْيُجْعَل اه ِلَگافرِينَ لی 











فیوضات رضویه (جِلم) ٣(٢‏ ك۷ تشریحات مدایه 
هي سيا 4ر۱) وَِپدًا لا تق حَهَادنَه عَليه وَلَأیکوارکان ء الگاور بت ا 
اه لانگاج علی زنیو الگافر اِقوئے تعالی <وَالَینَ رر بن بَعَضھُم زی : 


ورےگڑے 


َكِضِکر۲) وَِهٰذا تَقَلَ شَهَادَنَه عَليه َبُج,رِه بَتهْمَا العوَارت و۳) الایة رقم ٣ء‏ من سورۃالاتقال 





او کافرکسی ملمان نتر کان ےکاکوئی تق امیس ہے ا کی دم اللرتائیکا ریف مان ہے: اتال نے 
کافرو ںکومومنوں پ تر فکرن کات نی دی بجی وجہ ہے: ملران متخلاف ان لکافغ رک یگواہی قبو نیش ہوگی اود دہ ایک 
دوسرے کے دار ٹبھ یی نے ۔ جہاں ککاف راف ہے اے اپ ےکافر ےکا یا ںکردانےکا تصرف عاصل ہے ا کی 
ٹیل اڈ تھا یکا زیفربان ہے:'د ولیک جنہوں ‏ ےکقرکیاووایک دو رے کے نل ہیں“۔ بی وجہ ہے :ا لکافرکی دوسرےکافر کے 
زی می کوادیقبول ہوثی ہےاودان دوفول کے درمیان درا تکام چاری ہوتاے- 
شر 

وَلَنْبجْعَل الله لِلْكفرینَ غَلی الْمُوييْنَ سِا ۔((١)‏ الیۃرقم ٤٤١١‏ من سورۃ ام 
اوراللیکافرو ںکیسلمانوں پرکوگی راوتددر ےگا 

یف لاو کرای گے نت جس خاابآ ھی لاو نے ا ںآ یت سے چنال سی یں() 
7 کافرسلما نکادار یں )٣(‏ مکافرسلمان کے ال پر اشتبلاء پاػکرما کی ہکا 

(۳) کافرکاسلمان فلام کن ید نےکا ھکیس (۴) زی کٹ سلران گی زدکیا جا ۓےگا۔(جمل ) 
"ولف راہب وانے1 یں مین دوس تکہیں ہوسکتا۔ 

او پر مومنوں کےکارناے اوررفات وولا ی تکا کر ہوااب یہا ںکاف رو ںکی نہ تھی بین نر ٠‏ .00 ۱ 
سے دوسا زہکاٹ دیا۔ متدرک حا میس ہے رسول الڈص٥لی‏ الشعلی رفرماتے ہیں د ولف رہب وانے یس یس ایک دصسرے 
کے وار ٹیس ہو سک زسلما نکافرکادارٹ اور کا فلا نکاوارٹ بج رآ پ نے ایی تک عطاد تفر مائی۔ بای سمش 
بھی ہے سلمانکاغ رکا اورکاف مرا نکاوار ٹیب ن مکنا ہن وی روس ہے ولف جب وا ٹ ےآ پل مل ایک دوسرے کے : 
وار ےی ۔اے امام مرا رم الشعلییش نکچ ہیں۔ این جر مرش ہےکہایک سے ملمان ےآ پ نے عبدل اکم زقائم 
رکھنا زکاود یناہ بیت الڈ رش لی فکارق جکرناء رعضیان الس ارک کے روز ے دنا اور جب اود ہا ں شر کک 1 گکبھڑک ھتہ 
آ پکوا نکامقائل اوران سے برع رج کبکھنا۔ بی روایت مل ہے اومفصل ردایت مل جآ پفر مات یں شی را مسلمان 
سے رگا الذمہہوں جوشش کن می قھراز ہے ۔کیاددددفوں مگ ہ وق آٗ میس د متا ؟ ابوداووٹش ہےحضودسلی اوحلی یلم 

3ے کو اک 











ہے مم 





[ فیں ضات رضویه (ملام) 
فرماتے ہیں جومشرکگوں سے خلا ملا رھ ادر ان م رر ہے دہ انی جیما ہے این مردویہ ٹس ہے ائشد کے رسول رسولوں کے 
رجا عفر ت ویمصمفف صلی الیم فراتے ہیں جبامہارے لی د ہے جس کے دن اوراخلاقی ہےتم رضامند جال 
پیا می دے دارم نے ایا نکیا کک مز بروست تدفساد بر پا ہوا لوگوں نے دیاش تکیا کہ پا زسول لی ا علؤم 
ال اے دو ای شا اہ پ نے پچرفرااصبتنھارے پا کی ا یش کی طرف سے پا ا1 جس کے دن اور 
اخلاقی ےم ول ہو ال لکا ما حکردون با می ف مایا از یت کے ان الف کا مطلب ہہ ہ ےکا اگرقم نے شرکوں ےملمدرگی 
ایر نہکی اوران داروں سے دوستیاں ررش و ایک نتر ہا جا ےگا۔ ریا ضا یر ے مت دکھاۓگالوگیں میں ز بروست 
فمادبر پا ہوجاۓےگا۔ >2 
کافرکی لان یع ولامت ٹل اعاً 

علام راہن قد امہ رم ال تھا ی گج ژ ںکہ ایل ان لاق کافسلا رت1 اس بھی حالت میں د کٹل 
جن سکی۔_اودرابن من درم انتھای ےگ بی پان کیاےے.(انق×( 35677) 

اءاسلاب عقل ءیشن ول حائل ہونا جاپے سن طیوفت۔ول با ہوناچابے۔د رک میتی ول مردہون ضرددی ے 

علارکرا کا تفاقی ہےکہولی ہو کیاشروط یل اسلام ماوخت :اور کر +وناشرطے۔(یدایة المجتھد ( 2 7 12) 

ان 3ر ارم الڈرتا یک ہبیش کوناےے :سب علارکرام کے ہا لصرف مردگی وک بن سکتا ہے اوداس می مردہون ےکشرط 
ہے۔(اضیلا یقاس( 7/ 356) 

منددج یل شردم ٹم اشتلاف ہے۔ا ۔م یت ءلشنی دی صر فآ زادمردی ین سکتا ہے ۔ کراب ہکم کے بات می تکاشرط 
ہین احاف ا کی خاش کرتے ہیں تر ی تکیش رٹ علت ہہ ہےکہ :خلا مو اپآ پ پہوا یت ڑل اق لاد یک 
دوسرے پرود لیس ین کتا۔(مفی ای تام( 7/ 356) 

امام شی اوراام اتال نے ول کے عادل ہد ےکی شرطلگائی ہے ۔یہال پسلد سے نا ہرکی عدل مرادے قرط 
نیو سکرو ظا ہری اور ہنی دوفو لطور بر عادل )و٠‏ امش لی جا راس یش بہت قرع ادرشقت ہوگ :ادرفج رگا 
. کے پافل ہونےکاباعث من جا ےگا۔(کشاف القتاع( 3 ۸ 30) 

یہاں پرایک تح یکر ضرورٰدے :ہوک ہ ےکر گی قورت میں ریت رتا ہوا وی لہ ای کے ولی سے بن 
کرےاورال میں ان دوفو لکااختلاف ہوچائے جم کی ہنا اود و یکوالرام د ےک دہکتاب وسنت پرلھالنڈل رتا ایک 
بہت بیاخطر ناک متہکناء ہے ینک اس می کی مسلران پراڑی تہ ت لی جاری ہے جس سے دو دا الام سے گی مارح ہوتا 
ے۔ 


لن رای کال ت یقت پر دی ے پرامیانفئ رکتا لاج رح کےا قران انی شرب حدی کہا ات ہ ال 











فیوضات رضویه (لٹم) 
سے بن کیا جال ےکی اوراے کے سات ےی جا نکیا ا ۓےگااوداس کےیشجھا ت زال سیے جا میں گ ےلین اکردو انل کے باوج 
یلال ران سن کے باوج یی انا ارکرنے پراصرارکرےقودوکافر ہے۔ 
.اورایا شع مسلمان کورت کے نیا کاو نیس بن سکنا ا دہ ال کی جیب یکیوں نہ ہو ہک ای عالت بی اس ے 
ولایت اط موک را گورت ک ےق سلان مرکو جا نگی ۔فقہا ے ااف دمالک یکا موفن بھی ای طرع ہے جم رج 


صاحب رای نے یا نک/:یاے- 


عصا بات کےعلادودوسرۓ رش دازشمادیکرواسکتگں 


طرَلَیْر الْمَعَبَاتِ بن ارب رِلايَة ا2 
الْحَضَياتِ ء وَهہًا اسْیِحْسَا ء وَقَالَ مُعَتَّڈ ا 






تو و ہے 


وَهُو الْقَاسُ ء وَهُوَ رِوَاَة عَنْْ 
ٍى عَقة ول ابق فی ِكَ مُطْکرب وَالامْهَرُنََ تعَمَدِ : 





لكعَا مَ رَوَيْتَا 0ن الْرَِاَهَِنمَا مت صَنَالَقرَاَة عَن يَسنَّة عَيْر الْكفء لها زَالی 
لضبَاتِ اليْيَتَة َبیٰ عییقة ٌَ اه رب وَلَْكرَتَعقّق:الِبض إلی َن مر 
لمحت بالْقرَاتة الَايِكَة عَلی الشَقَقَ 

مرجم 


حصبات کےمطادو رق خی و ںای شاد کردا ےکی ایت حاملی ہے۔ ہیام الوغیفہ ےناد یک ہے ال 
کامفووم یہ ہے حصبر رش دارم جودنہرہوں اود اسان کی اھ رہے۔ ۰ 

ابا مئجرفرماتے ہیں زا یس ہے اریہ بات تا کے مطای ہے او می روایت امام ابوعی ےبھیمعقول ہے۔ائل 
ارے میں امام ابوٹپس فکاقول حفطرب (طورپرمنقول ہے زیاددشمپور نے سے زا نکی رائے ا مھ کے ساتھ ہے۔ان دولوں 
۵ کے جس ۔ا اوہ یی ہے :ولا یت ای بت بوئی ہے اکرش دار یکو 
خرکفوکی رف مفسو بکر نے سے جیا جا گے ۔اورعب ر 

امامابوضیف بیفر مات ہیں :ولا بر تظری ہاور نظ ( یی ضغنقت )ان لوکوں ىی طر فقوت کر نے ہے نف 
ہے جوائ یتر چا رش داد یکاما تک ہو جوشفقتکرنے پآ مادوکرٹی ے۔ 
ولا تع کا اتی وم 

ا جا ہونے یل شرط بی جک ہنا عورتکا ول اہ کا وی لکرے ؛ وک یکر بس الفدعلی ہل مکاف مان ہے ٭ وی 





ع ‏ غو 











[ فیرضات رضویه (یلہم) 
الاو کا ما یس ہوتا ہے ہے روک 
) می الا ص ریغ( ۲)7" 
جو بیتہ و وں ا سک با پ اور چا را کا دادا کل رگارت کا بنا امراس تا بین ہو نیا رکدر تک ما بتالی ءا رھبا پک طرف 
۱ سے بھائی :اور ران ہے بی کر جاور اکا ٹج با پک جانب سے چا نچ مرن ولی ہو * 
ِ علامہائن ای علیہال رح پک ہیں ۔ اکر یکادادان ہوقة ور سک بھائی وی ہوگاءاوراگ راک سے را بھا گی ہو ںان 
: مس سے ایک بھائی شاد کرد ےل ہے چاہددا شی سے بدا ہاگ خی کمد ا جاے 
رخ( وہر وو ) 
وو و ار ہت ۱ 
اییاب اور اون یا اس کے وی لکی جاب ےقول ہوگا بھائی کگا زی نے انی فطان “ک نکا آپ کے سات لا کیا او رآ پ 
دےقو لت ہو ےگہہیں :مس نے تج کیا ارول کی نے ہے موک لک فلان مم نکاغخلان کے سا تح کا حکیا. اور 
پکاویل کے :یش نے اپنے ففان مکل کے لیو لکی- 
: اورکخاف اما فٹ یقن لکی شر یس کے ہیں: نا کے پا ارکان ہیں جن می د بھی شال ہے اس کے افی رکا 
نہیں ہوتا ئن شون ویک انب سے اواکز او فی جات بے پان زان سن کی جوا مسا سے 
ایج ب دقو لکی ادا نگ بھی ہے.(شر یگیل( ر( ۱72 ) 
القتارغ یں درنخع ہے۔ایجاب وقول کے خی ایس ہوتاءاییاب وی با انس کے قائم مت مشلا کک ۰ 
الفاط ہیں۔اس لیے کیل مو جودگی کور تکا نا فارم پر سن اکر ناج ای نیس ۰ بلق شیا دی با اس کے وی لکی 
سے عتظدہون ضروری ے. کخاف القاع( 5 /۔(37). 
زاوکرنے والئے؟ تما اور حا مکاشاد کرد یا 


هو لا وَلیٗ لھا بَشیی الْعَمَبَةيِنْ جهَة الْقَرَاتة ات رع مولامَا اَی 
اَعْتَقَيا از لن یر الْعَصَبَاتِ ء وَاذَا غْيمَ اي فَلْرِلَاَةہلی ا لاقام 
و یی و گا کو مو رم مم کر جنپ ری 

وَالْخا کی لِقَوْلہ صلی الله عَليه وَسَلم طالسَلطانٔ وَلی مَنْ لا وَلی لو 


ھجم 
ج٘ سکاکوئی وی نہ ا اکوئی ایا حصہ نہ ؤجور شت دای کے موانے سے ہت جب اےآ زار نے والآ قاا کی شادگی ا 
کرد ےو ذرست ہوگا کیو دہ خری در ہ ےکا عصبرر شتے دارشار ہوگا۔لکان جب (لڑکی کے )وکیا موجود نہ ہو تو ولا ہت“ 


ا 


اسر ےی 











فیوضات رضویه (جلٹم) (4۲۳۸ 


حا دق کپ ردہوگی با کی دلمل نی اکر مکی ال علہیسلمکایفرمان ہے سلطان ا لکاوکی ہن کاو ول تم“ 
‌ 


گور ت کاو لی نہہواگ رق تی موق می حاکمکاناعب ہو وو گی شاو یکرپکا او رکف ردار ہاو لگران' کول یلام 
ہوی کی لوگ با ت مکی کر تے ہو ںتذعور کی اجازت سے دوشادییکردہگا۔( مموں الفتاوی( 32 /۔( 35) : 

اورائع امہ رجمرائڈ کے ہیں گور تکا ول یبھی نہ ہواو را نکھت امام اج سے م روک ہ ےکور تکی اجازت ے 
کوک اد لین ا سک شادیکردیا۔(پنی( 7ر( 82د ) 

)١(‏ بعضالجدیث اخرجه الشافعی فی "المسند“ ۱۱/۲ َاَعَغالیَ ”مسندہ“ ٦٦/٦‏ والدارمی فی 'سننہ“ 
۴۷۲ وابو داؤدفی ”سنہ“ برقم (۲۰۸۳) والترمڈی فی ”جامعہ“ برقم )۱١۰١(‏ وابن ماجه فی ”سنہ“ برقم 
(۱۸۷۹) وصحح ابن حبان کمافی الموارد برقم ٢۲ ١۸(‏ والحاکم فی ”لمستدرك“(٢۸/۲٦۱)‏ وقال 
صحیح علی شرط الشیخین۔ 
ولا یت لاب اسیا تی کا انا 

ولایت کا کے پاری اسباب ہیں لات بقرابت دار+ولا ءءماصت+وصایا۔ 

صحتہ نما کے لیے دی حشرط ہے او بھی عورت کے لے جا زی ںکرددولی بی خودتی ابا ا نکر نے ا فخیو ری سبب 
کے دی کے علاءکوئی اورا کا شیا حکرے ء نا اصمل می اورتہ قی قائم ما ماو رکیل ب نکر ہاو راگ رگورت تودتی میا ںکر یل 
یا ہاش لا ہوگا- 

ین مال کے باروش یہ جکیگودت جب عا قکراوزعدارادد با ہوقدہاپنے مال پہپودااختاررحتی ہےءاسےاس مل 
پوراتر نکر ےکاصقن حاصل ہے دو نل ط رر چا ے١‏ بس مس تو پاب جو کے تر فک کی ہے مناخ ید وفروشت پا چلرکرانے 
اور انا سارا با لکا پچھوتصصدقہ دعب وخ روکرکق ہے کی ای ککوھی اسے اس سےٹ کن کان حا نیس ؛اورضدت 
عورتکوا لکام کے لی کی اجازت درکارہے+ اہے دوکور تکنوارکی ہواوداپے پاپ کے ساتھدپقی ہو با خی باپ کے یھر 
برٹایشروں -- 

ارت کے لیے اتی اولا کے مالی می بھی تصر کر نے کاطن حاصل ہیی وا نیش ےکھاپ یی ہے :جی اکمرد 
کو تی عاصلی ح کرد ای ولا د کے مال می تر فکرسکماہے:اورای رع عورت اپ والد بن کے مالی سے جواس کے لیے 
با ہےکھ تی ہے اوداس میں تصر فکریگتی ہے ما ںکوا بے مچھو ٹے بچوں او نون کے ما کی ولایت حائل ہے :کیو دہ 
اپنی اوادپردوسروں سے زیاد شف تکرنے وائی ہے ۔حورت اپ اون کے مالی ‏ اون دکی اجازت کے غیرد تر فکرکق 

ہےاورتہای ا ےد ق یی ہے چا سے مادنا ےراشا ا چازت دے پالچ راد ت ادرف سے ہو لیا جائۓے۔ 


ہے ھتہ لے ہے 









فیوضات رضویه (بلرہم) 
عورت گی کت ہے جنب اس میں 
ہے دہ پچ کی مار ہو یاان سے اشی ہو 


تھی عاصل ہیک ہے۔ 


ٰ جب' پھر 
۱ ممتکےٹیہ سے 





تشریحات مدايه 
کاشردط پاکی جا یں اے ومیت کے ذر ہما لکی دلاخ تم تق ہے٠‏ 
بد ۔ثورت وف ما لکینگرا نکھی ب گی ےہ بل تطاقی دتف میں تصرف اورگرانی مس 


بغَيْييه ء وَِهٰڈ ےت لواَة لع مع ولائتہ .لت 
1 تَکَريَه کس ون اکر الوب لی مَنْ اَم برأیہ نَفَرَضَْۂ ای الاکد 
رَمْوَمْقَذ مُقَکم قَلی السُلطانِ كَمَا رڈ مات آ5 فرب ء وو رَوَّجَهَا عَيْثٗ مُوَفه میم 
َتَمْة اتی تَفُزْلْ لكَبْعَد ئِمۂ لْثَرَنَۃ رب ایر وَلفرب 
تَرنرلا ران تی اد عقد ا رآزرڈ 
تھے 
اور جبکوئی ق ری وی ا مرح سے غیرموجود وکا کے بارے می کو یعلم ہمہ بات چا ہ ےکراش وی کے 
ماب یش دوروالا ولیک یی شاد کردے۔امام زفرفرماتے ہیں :یا ئزڈیل ال کےقرہجی رش دارکی ولایت برق اررے 
1 ۔ ا لکاوجیے' :ال کک کے لے ٹابت ہوئی جک دوای ر مت دار ںکوکخوطار کے اورا کی خیرموجود کی و ے 
لایس ہوگی ۔ یی وجہ ہے :د وق رج موجودہواو گر ہیں سے ا کی اد کرد ےت درست وگ او را کی ولا یت کے 
ھراودور کر شتے دارکی ولا یت اب تن ہوگی۔ ۱ 
ہا د شیک ہہ ہے :یہ دای تنارکی ہے اور نظ( شفقت )ےمم لنزئیس ہےکراسے اکٹ کے روکیاجاف کٹل 
گیارائے ت اص نمی سکیا جاسکنا اس لی ہم نے اسے دو 
ہوا جی اک ہاگ رق رمجی ر شتے دارفت ہو جائ لیا ئی ہوتا- ۱ 
آووول‌ذیں ہے شادگیگ/+ ے چچہال د٤‏ موجود کال می شکمافعت ہے (س]نی مرح سے ) ا سںکیسلی چیک رمیا جا ےت 
بھم یں گے: دودٹی جودورکار ُ نے دا ےا لک رش داری دوری جے لیکن و11 سائی کے ساتحدقا مج ابی رکرسکا سے وووٹی جو 


روالےے رشن دار کے کپ ردکردیااوروددورکار شے دارسلطان پرمقدم 


...___''_ مم 








فیرضات رضویه (مٹم) تشریحات مدایہ 
خر یب کار شی دا ہے ال کے لئ صورت عال برخلاف سپاو ںکامرج ایک جی جیما ہو جا ےگا ادردوددنول برابر کے 
دکیشمارہوں گے اوران ٹس ے جواھی عق رک ےگادونافز ہو جا ےگا'اوراسے ستر وش سکیا جات ۓےگا۔ 
ش : 
خلام این عا بن شی لی الرح کھت یں 
ول ات ب صارغ وا ری لاب ہے پا چون ذ دی ابعدتی مکاح کادی ہے۔ولی گرا ح بھی ہو جائے اور ںاج 
گی نہ ےج بگھیلوڈکی:خلام کنیا کی ولا یت ا یکو سےا کےرشنہدارو یں ۔اوراگرلونڈ یآ زادوئی ادا یکاخ 
کوئی رم دوحصپہ ہے :نس نے اےآ ز.دیااورا کی ا بات سے لا ہوگاہدومرد:د ارت اور وگ الا رعام پآ زاریں 
مقدم ہے ۔کفو نے پیا مد باادردوۂ یش لکبھی دینے بر تار ہیتگرد اقرب اک یکا لحائ ال ےش کرت بگہ با جانا کرت ےڑز 
دلی ٹا ںکرسکتا .نبا اورنن اورونی فلام کے ئا کے لیے دی شرط ہے لیدلی ا نک لیا نیل ہیکت او روا 
عا لہ نے میرو یکفدے کا عکیا نو جیا نکچ ہوگیا او خیرکفد کیا ن ہوا اگ ہماع کے عراش ہوگیا۔ الہ ہاگ وٹی نے 
کو تکیا اورپ جواب نددباادرگورت کے پویجی چیداہوگیاق اب ا کا جا ۓگا۔ جس گور تکاکوکی حصبہنہہ :وہ اگ رانا 
اح جان بد ہوک ری رکفو ےکر ےق زکاب ہو جا گا_ جم کور تکو کی کےشو ہر نے تھان طلا ٹیش دے دمیں بح عرت ال نے 
انب وگ رٹیرکنو سے یا حکرلیاادردی راش یئ یا یکول سکاخیرکنو ہو معلو مت ڈوزت شو ہرال کے لیے عال :ول 
(رتا رءکتاب لاج ) 
نت او را ایت ےک۔سو نکی ال علی رآ لم نےفرایا می سےگگیا لگا کے لے ا لک اجازت 
جاےاگردہ خاش ر ہت ہیا لک رضامندی ہاوداگردوانکارکردےےقر ا پک ک یں ای باب می الو موی :اور 
ےی روایت ہے ۔ 
ام ناف رات ہیں عد یتال پری اشن ےپ اب لعل رفرماتے ہی ںک اگ ش رلک یکا ا کی ا جات کے افوا کردیا 
یہقف ہے یہا ںت کک رد با لغ ہوجاۓ پھر لکواخقیار ےک چا ہب قو لکرےاوراگر چا ہنشت کرو ےیئض نالتین 
ورك ھی بی قول ہے ملا رات ہی ںک شر لیکابلوفت سے پیل یا رئنیس اورندجی کا انقیار نا جا __ 





حضرتسفیان ری ءامام انی اود دوس رے ملا رکا می قول ہےامام‌اجمہ اوراخخا یکچہ ہی ںک اکرش مل یکا وسالیظر 
لا لکی رض مندگی مے ایا عکیاگیا و جال کے بعد ںکوکوئیا تار اق ٹیس رہتا۔ا نک دیل حخرت ماککی حد یٹ جک 
یک مکی الف علیہ د لہ یلم نے ان کے ات ھفوسا لکی عم رم شب زفافگذاری حضرت عائحتیفر ال مہی ںکہ کر کیج 
نو سال ہوقدول جوان ہے ۔( اح ترذی: جلداول:عد یفنم 1109) 


فیوضات رضویه (باشث) 





علامہائکن قد امہ دص الش رکچ إں- 
وی کےلضی راب یں ا ددرت اپےتکاح خود ماک ئیس ہے؛اور( و کےبغیر) نج یکو اورا سک نیا ح۲ 


سے اورگور تکا ا عکرنے مادص ر کول جا ےا صرفد لال ہر دی جاسکا نہ ووخوو 
اپ شیا ح کےا ا لںکا فا یس ہوا ۔ھ(اخ این تا( 8(7) 


کی نل ٹکرک فی لمکا دن زی فربان سے ٭ ول کےاخیرنکا نیس ے۔ 


۱ (سنابوداووعد یہر( 2085 ) ملح زی مد ٹن( 1101) 
غیت حتطحہ ک ےگ کا ین 
(وَالْعَيية لقع اك یتو لت لھا اویل فی السَنةزل تر زَا(ةة4 
وَمُو اخْیبَارُ القدُورِي .رَقْلَ آذنلی مُڈو السَقَرِنَه ا ِيَاتَۃَفُصَة وَهُوَاخَْتازبَْضِ. 
الْمُتََحْرِينَ رَقِْل زَإِدا کا ات بف 002 اي ء رھدا 
رب ای اْيقْيِلَتَه لا نکر یناہ رآ اید 000 ۱ 
رس 
یہاں استدال ہونے وانےئو یہ تفع سے مرادیہ ہے:دوق حیرشت دارایےیشھ رس قیام پذ ہو جہاں سال شش 
صرف ایک مرج ہوا نے کے نہوں۔امام ودرک نے اسے ہی اخقیارکیا ہے .ایک قول کے مطالق اس سے مرا و نف رک یکم تین ز 
رت ے کیوکسف رک یکو یبھی انچ یں ہوتی یج سا خی نبھی ای بات کے قائل ہیں ۔ ایک تو کے مطابی ال سےمرادبی 
ے :ا کی حائت ای ہوک کی را لم ہون ےج ککفدکے اتد سے لے جانےکااند یہ بیدا فقہ کے یاداقرجب ٍ 
ۓے کیکگہاصورت یں ال کی دا یت بائی رکٹ می شفق تکا ہو پا یں جاۓگا- 
یہت محتطعہ کے اظظہارکا یان 
علامہابن عاہد بین شا ٹی شی علیہ ال رح لیت ہی کہ ذ تیرہش کہا ہےکہائمع یہ ہ ےک کرای صورت ہوک حا رکقوہ ا کی 
. اتفاراورا کی راۓ معلو مک ن کیک اوت ہو ہے کاخطر ہو یی تفہ ہو او تاب ایصورتگ 
رف اشاردے۔بحر میں مجعینی اوسویے سے نقول ےک بی اس سے اور نہایٹش ےکر کوا اکر شا نے اخیار 
کیا اودائمیپشل نے ا کٹ کی ہے اود پرایرٹش ےکی اتربفق ہے اور م سکیا کہ سفق کے اشہہ اور یک اکٹ 
ماخ رین او رکٹ متا ری کوئی تھا یی ہے 
اورولی اقررب غاب ہےاس وقت ور دانے وٹی نے کاب کر دیا تو و ہے اوراکرا کی موجودگی میں نکا ح۴ یا اںکی 


س۔..___'_ مم 


فیوضات رضویه (ملاٹم) (4۳۲ : 
۹ اپازت ہقرف پل ا کاسکو تکاس برا الال ا جاز تک شردرت ہے یہا ںت کک کرد اقرب کا میں 
م مد ہو گی اجاز یل او گر ول اقرب نے اجازت دی نہدکیاودمرگیایاطاب ہوگ کراب دلا متا یزور 
ٰ والےےد کی3 ا لک ا کرد نا جا یل کراب ا لک چریدا جازت:رکارے۔ 
دوک اب ہونے سے رای ےک گر کاتفازکاجا داش نے پیا میا ےا وروی ہے تھے پا 
رک کرد قرب فقو رام یدک وکا کاچ مل نیدلا یشرش چپ اگل کا کبل 
ملومکیس اورولی ایعر نے فا حکردیااوردواب ما پرہوان زوا ُا ویا۔(ر ار کناب اکا) 
اک انا نز دی کت برفلی کانے سےئو ح1 
شۃک یور کون ہوک یا کا شویرمظل ٹکیا اکر دودفا تک عدت ؛ش کی مقدارا ام طلاق من بتائی ہے 
ارک پھشادکرے ودازاں اکا پیٹ رس رسے دائ لآ جا ےتا کے لے بی ہے“ کر دہ دوس رے و ہے پرا 
جائے ادددہ پش برپر ال ہوگ ین اگردوسرے شوہرنے اس سے میامعتکی بل رت پعر لزا ضرودگی ہے اور 
دوس رے تو ہر پیر ودک ےک١‏ اشک یاگورقوں کے ہر کے مطاق اسےہبراداکر ےلان مرت کے ز مان کا اھ ددم ےت ہ رکے 
ےئل ہے۔(ا ما یں لاح کےا ام ؛مل۶ع۵۲٥)‏ 
عورت کے اپ اور ۴یس کون کا حکروا ےگا ؟ 
گا اَم فی المَخْْنَة ار ری رن 
ری يرْمُت : رفا تعكَة ڑم ون از 
الَْْمفی ارت . زطزو ا ِلوا تین یی 
تم 
اوربجب اوت شاوک شال کااپا دی ںہ جو 7 س2۷ کردا نے بی ا کاو ا کابڑا 
ب ےگا یمام ااوعیقراورامام ابو ایس کا وی ہے۔ ا ٹر مات یں :ا لکاباپ ہی ے۷“ یراس مس اس کے نے سےزیادہ 
حقتہہو ے۔ ان دنو ضر یر سے :مھ ہدنے مر بناعظدم اد یدلایت اکپ پا ارے ہل 


یا شفقت کا نار ںکیا جا ےگا جی کہ انح بد ددوں کہ توم تد لی پیم ہیاس )اق بز 
تعال یبر جاتاے_ 


















فیوضات رضویه (جلاٹم) (۳۴ ۳پ 

جیورت کےاولیاء تن لف مل ہنا حکرایا 
طرتکردگ طب ےردامت ےکوصول اگ اي ؟؟ کے فرا جم یںکورت کے دوولیوں نے ا ںکادو 
لہ ریا حکردیاقدوالندوفول شس سے پیلک یگ ہوگی ورای طر اکرکوئی شنل ایک کرد دیوں کے ہتفر وشتکرے 
7 نون ےکی وگ ۔یدیڈ کن ‌ے- 

الم مکااس پل ہے ان لعل مکا ا نی کوٹ اخ نپ سک راگ سی قورت کے دووی ہوں اور ایک اکا شیا حکزد ےت 
دو پیل دال ےک تیدگی ہی ادرددراحائ ال ہےاوراگرددنوں ایک ہی وت یں ڈیا عکز یتو دنو لکاحی با ہدک سفیان ورگ 
اور راوراسحا یکائیقولل ہے۔(جائع ترجری: جلداول:عد یٹم 1110) 

حعقر تر کی ہی ںکہرسو لکریمملی الف علیہ یلم نے فر بک ورت کے دووف ال لکا یا کرد دشورت التا 
دونوں یس ےا کے لئے ےجس کے ساتم شا پیل ہواہے اود یش کسی ایک چیک ) دداآ دمیوں کے پاتھ یت دہ رات 

کسی عورت کے دووی ہو اوردوٰوں و ا ںکورتکا شیا انگ ا نک وقں یش دومردوں سے دو یں بای طو رک پیل ایک 
ولن ےم یہ۲شھ یس یکا عکردیا پگردوسرےولی نےکسی دوسر نس سے یا ئکردیا تو دوصرے ول یکاکیا ہوا کا ہ١ل‏ ہوگاادردہ 
عورت ائیأٹف کی بیو ہوگیاجس سے پیل کا ہوا ےن رگم صورت یش ہے ج بکدوفو ول ایک ہی دج کے ہوں 
نی دونو و ںیسا تق رایت کت ہوں۔ 

اگمردوفوں وی ایک در ہے کے نہ ہہوں فو پچرددوٹی متقدم گا جواقرب ہوسش یق می قرابت رتا ہولہز اائل صورت مل دہ 
عورت ا شف شکی بوئی وگ جن نے اس کےےت رح قرابت وانے وک نے ما ںکیا ہے چاہے اک نے ےکا کیا ہاور ہے 
بی لکیاہو۔اوراگرگورت کےکیاں درجدانے دوولی ا لک کا ایک وقت میں دوا نگ الک مردوں سےکردیں ملا یک وی 
نے زی ےےثحا کیا ایک ائی وت دوسرے ولی نےبکرسے ا لکا میا کیا تا فصورت می فقطور رام فلا ءکا سکب 
ہےکردوٰوں دی کا باٹل ہو گھ۔ 
جب برابردرہۓ وا نے دو ولیؤں ے وواشنا ا کیےٹاں مکردیا 

علا علا واللد ہنی علی ال رح گلھت ہیں ۔ ایک در کے دووٹی نے بیک وت دچنصوں ے ایا حکر دی اوردفو ںی خج راک 


دوفوں بیس سے اس کے لے سے یے پل بے( تی ابود اد ضمائی داری ) 


ساتح می عورتں نے سور کیا .اذ ددخوں موقوف ہیں اہ قول انل سے ج سآ ای کو چائکرے جائز سے اوردوسراضل اور 


دوٹو کو جات وکاڈ دونوں ہل اوردونوں نے ان ماڈیااوزقورت نے سو تکیانو جو یکا حکردے دہ ہوگا- 
اورا کروی نے وا کردا عور ےک کپ اس نے سو تکیلگراس دنت شوہرمرچکا او یا لینں اوراگرشو ہرک مر 











فیوضات رضویه (لثم) 

جانے کے بعدکبق ہ ےکمرمیرے اذان سے مہرے پاپ نے ای سے نکا ںکیا ار کے فا0 رت قول) 
جاۓگا پاارٹ ہوگی اورمة ت واجب ۔اوراگرگورت نے ییبیا نکیا یاکرمیرےاذن کے اضی رثا بالگ جب نیا کی ری 
مر نے کا کا کی تاب در کول مر اب نہ ریا ےگ نٹیراٹ سر ح حر 
ہے اعذ تگزادرے ور نی ںیگ ٹیا کر چا ہق و ت کک روک جاۓے کب انےاچا کا.ا ہداعا نکیا اب بر 
عم تکیون رکا حر ےکی ۔(ہ درفتار تاب الکاع) : 

حلاص داہن عابر بین شا بی لی علی ال رح کھت یں۔ 

توبیاوردرشش ہو اقر بکی خی رحاضریی میس ول ابع رکنیا کااخقیار ہے اگرولی تقر بک موجودگی جس ول ابعدرنے 
کا د یت ید اقر بکی اجازت پر موقوف ہوگا: خر عاضنرکی یہ ےکس اھت 4یا ات بعد پر وک گی والا دای ا ے 
جواب دا جازتکااتظارہ شدگرتا ہواددای خی ہے-۔(رفتا رکاپ الكاع) 











ْ۶ 
کنوی 22 ای مطایقتکامیان ۱ 
: مصنف علیہ الرجمہ نے ال سے پیل اویا راکفا کال باب ذکرکیا ہے فا ت کے ابا رم کوئی شی یس ہے۔لبذاکتو 
ہون ےکی صورت ئ جب و غیرکندے ہیا حکون کرنےکا تق رکتا ہف ہا کت جس خابت ہوگیاہے ۔ول یکپ ای 
یو تق کے پش لآظصنف نے ایک تن نل یا نکردی ہے حاکرکفوادرخیرکفوکااتیازکرتے ہو ئے کا کے اولیا اپے تق 
کو ط ریت سے استعا لکرییں۔ 
رفص کہ اب الاکغا کے بعد ذک رن ےکی دوسری وج ہوا ےکر اس میں مکل وی ہوں گے چوک تلق ہوں سے 
ج نکی ہفیاد رکفو فیادبرنکا ںکرنے انکر نے کے ا ام ةابت ہوں گے۔ 
فیا می کن کے ایا رکایان - 
'. جنکتۃآ بی ایك نکرلھ فان صلی الل علِ وَعلَم (لاا برغ يّت 
ا زایاغ ء وَلَيرَرَجنَ ال بن الَكقَاو را رن ایام الْمَصَاج بَيْنَالمَتكاوَْْنٍ عا 
جَايهَا :لن الزَرْجَ مُستفرش فلا تَفیظّۂُ قَنَاءَةالْْرَاش ۱ 


ہم 


وو ا 
".جا می کڈ وکا تا کیا ا ے اٹ اکرم صلی حیلم نے ارشاوف با سے وا نکی شادی ضرف ان کے رپہست 
کر اودا نکی شادی صرف ان کےہم پایاوگوں ےکی جاے“'۔ا کی مل ییہے۔ عا مود ہمصارغ پم اوک کے درمیات 
یک رت ہیں ۔ا ک ورای ہے :کی بڑے خاندا نود تکس یکرحیثیت رک دا یٹ کے پھل وم لیے می ای 
کی یی نے نے انثا رککی ہے تاس ل ےک اتکی ا ۓےگا لی نئورت کےہم پلہدنےکاع اس کے پرخلاف ہا 
گیاوجہیہ ہے :شو ہر نے اسےاپنافرائش بنایا سے ففراش کا کت رہونا ا ےففہناً اک ئی کر ےگا- 

)١(‏ ارجنہ الدارقطنی (۳۹۲/۲) والبیھقی فی ”السنن“ )۱۳٣/۷(‏ وقال الدار قطنی فیه مبشر بن عبید متروك الحدیث احادیتہ لایتابع عابھا۔ 


شا کےکٹویس اتفاق اہب از 


سے۔___ مم 








فیوضات رضویه (ملیئم) 
حضرت ما تفر الی ہی ںکررسول ایک اش علی رآ اہول نےف ایاپ نیلفوں کے لے (ا ئن ی ورٹو ںکا) اتا بگرواور 
کھوڑوروں سے کا حکرواورکغومرد دویں کے نا می دو( من این ماجہ: جلردوم :عد یٹلم 125) 
تس مقار توف اور وڈوں ے عابت ہے تھیلات ےط بجائے خود گاج ئل کھت ہونے ہ 
اضارباقاقے۔ ۱ 
اس مت کا اخ متعدداحادیث ژں۔شلالاتدکحوا النساء الا الاکفاء ( دارقطنی ء بیھقی ) 
تودق کی شادیاں نکر وگ رن لوگوں کے اھ ہوکنوہوں یا علی ٹلاث لا توخرھا ۔الصلوۃ اذا ات ء والجنازۃ 
اذا حضرت والا یم اذا وجدت کفا ( ترنریءعاکم(ا ےی (رشی ابع ) !ا شھنکام ہیں جنکوفال نان یاپے ایک از ٠‏ 
۱ ج بک ہا لکاوقت ا جاے ہدوسرے جناز وج بک ہت رہ جا ہق ہہرے بن بای عورتکا اح ج بکہ ال کے لکتول 
جاۓ .تخیروا لنطفکم و انکحوا الاکفاء : 
7 پیل داز نے کے لے اٹ یکورں اش سکرداوراپٹی گورقوں کے کاب ا لے لوگیں س ےکروجوان کےکفوہوں ( ہے 
حد بث حعفرت ع کش (رنی الٹرکنہا) انس (رشی اشعد) پھربجن افاطب(رشی الع ) سے لد( رقوں سے مردی ے۔ 
اھر ان ےکتاب لا ارم جعفر تی 2ری العن) ما زیو لوا لکیاے:یا مسسعسن فسروج ذوات 
ا الأحساب الامن الاکفاء ۳ ۱ 
میں ش ری پگ ران ںکیخورقوں کے کا حکخو کے وا می او تر نے دوںگا۔ یت ےا کی رٹیل رد مق مل 
تل کاص رم قاضای جک یڑک کے رکش دیتةوقت بد ھا جا ےکردہشھی اک جو کے یں ۹اگرجوڑ 
کانہ+وق یا شی لک جا یکہان دوفو ںکاباوہو یگ 
(۱ممکفو(برارکی) می اپارس کا ۹گ کو( ارگی) کا اقب رصرف مردکاطرف سے ہبی عردورت ک ےکخ میس 
بنا چا گور تاگرمرد کےکفوم ہو کول میں اورااۓ لاحم کات ہوگاع م سکن تم ہو چا ےق گگھ 
مرن یس چی ریس میا کے وت برہیزگا ادہش بدکارہوکی تق کان وگال 
فلا بد من اعتاربالزفاء ة من جانب الرجلء لا من جانب المرأۃ: لان الزوچ لا پائر 
ہرمبعلم الکفاء -ة عادة ۔(الفقہ الاسلامی وادلتہ رای جمھور الفقھاء منھم المذاھب 
: الأریعق. 7 ۱ 
( فامت کے لیبن اورد ات کے علاو کی اور زج زیادەشدتنئشس بدلی جا گی اکی ےک ہاسلام می صب 
فس 7نا الہ ال ددوات اود پیٹر وی ہویش ہے ہراچ عارتھ یں اداملل چیزد ین اوت ی ے(ان 





سے 











تام وں می سکخواز دواتی زنر یکوخوشگوار بنانے کے لے بی نظ رک کیا لکن ضروری را ازںد گیا۔ 
فآت یس چ چچززوں کے اعقبارکابیان 
کفذادت یل بے یزرو ںکا انار ے :ا نسب ڈااسلامء ۳مف :تہ ۵دیانت: ٦‏ مال۔ 
ریش میس سیت خاندان ہیں دوسب با مکغو ہیںہ یہاں نج ککرترشی خیر پشی اش یاکفو ہے اورکوئی خی قش لی کا لن 
ٹیں قرلیٹ کےعلاد ور بک ا قوش ایک دصر کیک ہیں ءانصار مہا جن سب ا میں برای ہیں نی انس لع یکاکخو 
نی گرم :- لی نک اک شراضتن بک شرافت بذق تلق ے- 
جوخوزسلرائن ہوا]شی انس کے باپ دادامسل ران نہ ت وہ کا یٹس جن سکا اپ مسلران ہواو رش کا صرف پاپ سلمان 
ہواںپکفس ج سکا وادائی مسلران ہواور پاپ دادادو پشت سے اسلام ہوتذ اب دوسری طرة فا چزیادوپں سےاسلام ہ٭ 
کفوہیںگر پاپ دادا کےاسلا مکااخقیارخی رب میں ہے +عرلی کے یی خوجیسلمان ہہوایاباپ : داداسے اسلام چلاآ جا ہوسب بدابھ 
ہیں۔( غاب درفتار) 
عد مکفامت کے باوج رفا 
ام آیک اہم سن ہکذا مت کا ہے ۔یکغا مت کتملق جنیادی طود یرف سے ہے ۔عرف م لپ چو ںکوساتی اقبار 
سے اور کا سبب مان لیا جا جا ہے ۔ گر اولیاءذ مرولا یت لک یکا رشند نچ چجھے جانے وانےلڑ کے س ےکرو ری تذ بیلڑکی کے لی 
اعت مار ہوتاہے اوراگ شیا حکرنے والا وی پاپ یا دادان ہوق ا ںکومطالتف کا حاصصل ہےءاسی ط رح اگرخود کی اپنارشد 
اپنے ےن سکلڑکے ےکر تےق یہ بات ا کے اولیا کے بھی باعث عا تھی لی ہے بش نعرف چو ںک رات ریو ٠‏ 
یز ہے؛ااس لی ےکفات کے معیارا بھی بد لن مر ہے ہیں ۔چحش دفعالی بھی ہوتا ‏ ےکیلڑکی رشتے کےاتاب کے لیےےی 
اورمعیا کت دی ہے۔خلا :ایک لڑکا خاندان کے اقبار س ےکم ت کچھ جا اہو لین اس نے اعل ینیم حا کی ہواورمجاشی 
ابا ےبھی دوبہت و ریش میں ہوق لح کیا لی اورسای معیارکوخاندان پت بد ہیں رٹیل اگ ری خودایارش نکر نے 
جویرکفومیس ہوق اح مضعقد ہد جا ےگا ال۹ 
اس سے یس حنپ کے یہاں دوقول ہیں + ایک بک مکاح معقدہو جا ۓےگا :لن و یکواس پرا تر ائ کر نے اوراشی سے 
رق ا٤کرمے‏ وب کرنےے ک۷ اخقیار ہوگا۔ بی ظاہرروامت ہے اورعام طور یرف اہرروابیت پدیاچاتا ہے لیکن متاخ رین 
اتا کی راۓ بی ےک رای زیاح مضعقردینیس ہوگااوربعد کےفقہاء نے ای پر فی ادیاے۔ 
مم جوددصودت عالی یہ ےک یسے جیےلاکیوں م رٹل مکی شر ہہ دی ہےہ دہ لاح ہس اپن فی اتا رکاستوا لکرا 
جا تی ہیں او لیم رستاخی معیارادر ما عکی م7 پگ یکودودوسرتی بات برق پگا دق ہیں۔اس ل ےنت اوقات اولاک معیار کے 


ہے[ _۔ ے۲۱۔ ہے می ہمہ۔ 








فیوضات رضویه (صلنم) ٍ ۱ تشریحات هدایه 
اط سے یرکف یس نکا عک رلیقی ہیں ء او کواگرچریرشتعد کا تک وجرسے پیندٹل ہوتا بن جب نا ہد جات ودال 
راس ہوچانے می ہی ای عز تکاجف لئ سؤ لکرتے ہیں ۔ اب اگر متاخ بین کےفۃب یکوکیاجاۓ و اع نیس ہوااوران 
کیازندگ سیب تک زنک قراربال ے- 
یذ ااگر یلکن اورلڑ کیو ںکاپے رشتول کے انتاب می اولاکیا رات ۓےکواہمیت دی چابے :لن اکر ھا لہ بالقہنمانزن 
نے فیرکفو یس ول یکی رضا مندکی کے بخیرنکاح لال یا شرع مہو جا ۓےگاذالہتراولیا ای کے یہاں مراف کات عانصل 


ہوگا ۔ اکر اولیاال مارآ پر امو ہو جانی ٹبیا نانذرےگا۔ 
خی کیو یش کا کر نے وا یکورتکابیان 
ط21 زُجۓ الْمَرَكه نقْسَیا بن عَْر تُفْزِيادياِ ان 
الَْارِ عَنْ اَفيهِمْ 
رم 
آگرکوئی عورت یکو می شادیق یی جے ال کے اولیاءکو ین حاصل ہوا جس وک کے درا یگ اکروادیی 
کاپ ذا کرای ہونے والے عارکودورکیگیں۔ 


غیرکفے جس ہونے وا ل ےنا مس ف ہت یکی الا روایات 

اگرعاظہ بالذد لکی !بات کےافیرخیرکفویں وکا مک لے ال کے جوازاورعد م جواز سس 
انعقا کے بارے میں ات احاف سے دو مکی روایا تۂمقول ہژں_ 

اما فک فا ہرالرولیۃ کے مطابق ا صسودت ئل (چوکدڈوں عائل دا یں ار جار طبر ٹر ڈو ںک پر 
کرت ہوۓ نیا عکیاہے ) نام منعقد ہو جات ۓےگا۔ ال ہت وٹ یکواختزا ا کات ہدگاوددہ چا ا عدات کے ذربیے ا ہاگ 
2 کراکتاے۔ 

(:احا فک را ہرال رولت یہ ہ ےکرالما نیا صرے سے طحق جیڑیس ہوگا ال پاْا ماب لاگودہیں گےاورشران 
ا کرنے دلوں یں ےکی بتز مائرہوں گےےان دوفو ںکواپئی م تی سے دوس رک حکہ دش کر ن ےکی اجازت ہو مناخ یی 

فتہائیں ے؟کٹرنے ۶ را ہرالرولیۃ برغ کی دی ےج یج دوس رے فقہاء نے نامرا لروایۃ یرف کی دیا ےا ضاف ےردووں 2 
کے فی وی نول یں-۔ 

ایم لہ واخلاف مو یر بد ۃ کے مطال ق کی علت اور ہےاورقی را . 


کےہابق ای مل اورے۔ : 1 
وت وھ رج 








قوا نما کَفعَا لضَرَرِ 


5 











ما ہرالروایت کے مطاب فک کی عللت بی ےک دوفو عاگل دبا ہیں دوسرے بیکہانکوشیت انسان اپنے مال اوداپچی 
زات می ولا یت کا ارح ال ہے اودرانہول نے انعقا را کی میادی شرائکا(ایجاب وقول ) کوگواہوں کے سا نے استعال 
کیاےلہذ انا فو مق ہو جا گال تگورت نے شرئی اور قاط سے وبدب ینحاطیو لکاا ا بکیاے- 

(۱ نے نیا کے لے فی شرتیطریقہاستعا کیا ےشن دی کے تسا اورسریستی یل ذکا نی لکیا ےک خی مہف باشاور 
رم فطریڈدے۔ 

()دوسریٹٹی یک یروش ائی نے نا کیا نجس سے خانالی ردسے و لی زی اود تھی ہوئی ے۔ہدا 
اس لان کے واسیلے و یلو ہ اکسا ما کے بار وش سو ہپ اورفورکرے۔ 

اگمرووٹور پگ کے بعداس تھے بے پناک چوکہ با یرش ری حطر یتدے ہواہے اودال مل ای کگونہ عاری ےئ زی بی 
ہوئی ہے اس لے رکا ں نکی ہونا ان تق دی بز ری عدالت لڑ کے کے خی رکفو ہون ےکےدوگواہوں سے اب تکرکے میا تن 
کرسکنا ہے جن حعرات نے خی رما ہرالردایۃ کے مطابق فق کی دیا ے ا نکوصوی اورردایات سے عا مہو بالغعور تکونکاٌ کا 
افقیارعلہم ہوا ہے انہوں نے ان سب نو دردایا تکیسلیمگرتے ہد بے زیانے کے ھا تکی جتاء بس دللیاب عم 
انعقادژحاح کافذ کی دیا ہے اوردوحعالات ہہ می سک بت سے وٹ ای ہیں جوعدرالت اورائس کےطر یقکیار سے ناداتف ہیں ہذا 
2 ثیاح کے معاملہکوقر درک قراردیا جا فو ال سے بہت بڑگ دشوارگ اود پ یقالٰ ہو فیصیھی یں ہوگا حالا ت نرہ 
کی مناء رد وعدم انعقادثامپ کی د نے ہیں تکیثودق ںکی جاحب سے رکفو نا کا سلسلشتم ہو جا ان دوفو روایات 
پ ماما احاف کے ناو مو جودہیں۔للا فیا مدکی شی خان می ہے 

اذا زڑجت المرأة نفسھاغیر کفوء کان للاولیاء من العصبة حق الفسخ ولایکون الفسخ لعدم الکفاء ٠‏ 
ىة الا عند اللقاضی لانہ مجتھد فیە ‏ وکل واحد من الخصمین یتمسك بنوع دلیل وبقول عالم فلاتنقطع 
الخصومة !لا بفصل من لە ولایة علیھما کالفسخ بخیار البلوغ والود بالعیب بعد القب (فتاوی قاضیخان 

علی هامڈن الھىدیة) : 

ادا وئی الشکی ری یس ہے۔ 

شمألمرلة اذازوجت نفسھا من غیر کفو صح النکاح فی ظاہر الروایةعن ابی حنیفوھو قول ابی 
یوسف آخرا وقول محمد آخرا ایضا حمی ان قہل الدفریق یثبت فيه حکم الطلاق والظھار والایلاء 
والیپارٹ وغیر ذلك ولکن للاولیاء حق الاعتراض ۔ وروی الحسن عن ابیٴ'حنیفةءان النکاح لاینعقد وبە 
اخذ کئیر من مشائخنا رحےھم الله کذافی المحیط والمختار فی زماننا للفتوی روایة الحسن-۔ وقال 
الشیخ الامام شمس الائمة السرمخسی ۔ 1 


سے.۔'''_ مم ارہ 








فیوضات رضویه (یلش ۲ ۱ 

روایة الحسن اقرب الی الأاجتیاط کذا فی فاوی قاضیخان فی فصل شرائط النکاح <وفی ' 
البزازیةڈکر برھان الائمة :ان الفعوی فی جواز النکاح بکرا کانت او ٹیبا علی قول الامام اعظم وھذا اف 
کان لھا ولی فان لم یکن صح النکاح اتفاقا کذا في النھر الفائق ولایکون التفریق بذلك الاعند القاضی 

۱ اما بدون فسخ القاضی فلاینفےخ النکاح بینھما وتکون ھذہ فرقة بغیر طل (فتاویٰ عالمگیری) 

گرجن عالا تم مخاںن نے خی نا ہرالر ولیۃ کے مطابق فی دیا سے وم وجودوزمانے ناف تے اب و عدالت کے 
مر یقکار سے نضیرفلکی کے اولیاء واتف ہیں بخودلرکیاں عدالت میں چاکر نا عک لق می ںہ اخ یرکن ہس فا ہن ےکی 
صصورت ٹل اولیا لگ راس ملا پر دای نہوں تی بز رلیبعدالت نا تن کرانے می کوئی دشوارکی نیس ہو الام ت؟ ال 
سےلڑ کے کے غیرکنوہوں ۓےکوخایر کرکے خاع جن رایت ہیں اس لی نکی ما ہرال رو کے مطابق دیا جانا ہے۔ اس طرح 
مت خی نفنتہاۓ احاف ٹیش بج یہن نے مھا ہرالر وا یۃ کے مطاِق فق کی دیاے 

)١(‏ ھا قلہو پا کا تر فعق نا نعسویس ق ری کے مطابی لہ انا ںکوناف او رمعقرقرارنرد ہے می فص لک الف 

: ہولئ۔ 

(۳)اضاف کے متون ار یش ای ما ہرالر وا کو ختیا کی ایا ق نی بات کنا نیا کے لئے عدالت جانادلی ے 
لئ ایک تل ضرر ےن ڈیا کو بل قراردیے یں اس سے (یادوضرر ہے مل :خی رکفویشس جھ عا ہد بالغگورتل بدوں 
اجازتدول نیا کر ہیں اکٹ وبتتزان جووہی مس مک ہا تقر اردیا جاۓے زا 
کے تیج مس ان کےتعلقا تکونا جا ئکزاورز گناہ ےگا ساس میس ذزیاددبضرز ہے انی وجہ سے صاحب بدا لان ےککھا ہے۔ 

فی انفاذ النکاح وان کان ضرا للالیاء وفی عدم الانفاذ اکبر ضرراً 

کن امورمی ںکخواور برابر یور ھا جاۓ گا جانا چای کشر عت میں جشطر عکخودبرا ریم شتصب ونس بکاانتپارکیا 
اہ اس طرع دیات می لپھ یکفوکااتتبارکیا جا ۓےگا]شقی دیدا حور تکاکفودیندارمرد ہے فاسک دفا رآ دی ان ویش ہے 
خرن بکیثورت اوراش کے نادان میس ج٘س قد ردیاخت اود دیندارگی ہوگی مرداوراس کے نمانلدان می بھی اس قیرددیندار یکا 
دیکھاجا ۓگا اک دوفوں یہ م1 ہی اورموافقت پیر ووزناختل فپ پیرا+وگا عدمموافش تک وج سے رشن برقر ایس روک گا 
اہر ےکیعورت جب دیفدار ہوگی قے وہ پل دی نکی بفیاد پےکرنا اہ ےگی شوہ راگ دیفدارنہ ہو فسق وفاجھ ہوق وہ پل مل 
ا ہروا یکامظا ہرہکرےگاجنس سے اختلاف پیا ہون اہر ہے اس لئ ش بجعت ن کہا ا سے پل رہ دی دیٹدار یکو دیھا 
جاۓگا۔ : 

اعلم انە قال فی البحر :وقع لی تردد فیما اذا کانت صالحة دون ابیھاٴاو کان ابوھا صالحاً دونھا ھل 
یکون الفاسق کفوالھا اولا :فظاھر ھا کلام الشارحین ان الغیرۃ لصلاح ابیھا وحدھا فانھم'قالوا لایکون 





00 007ا 





فیوضات رضویه (ِلمم) 





الفاسق کفوا لبنت الصالحین واعتبر فی المجمع صلاحھا فقال :فلایکون الفاسق کفوا للصالحة ۔وفی 
الخانیه :لایکون الفاسق کفوا للصالحة بنت الصالحین فاعتبر صلاح الکل ولم ارہ صریحاً ۔ (فتاویٰ 
شامی کتاب النکاح باب الکفاق 7 
وفی الھندیة :کتاب النکاح .الکفاء ة تعتبر فی اشیاء (ومٹھا الدیائق)تعتبر الکفاء ة فی الدیانة ڑھو 
قول ابی حنیفة وابی یوسف والصحیح کذا فی الھندیة فلایکون الفاسق کفوا للصالحة کذا فی المجمع 
سواء کان معلن الفسق او لم یکن کذا فی المحیط ۔ پھر کفاء ت فی الدیانة زیادة دن ونقصانر 
دی نکاچی شررانے افقبارکیاہعورت اگ رم زمانے سےساران ہے فوسلم مردا انوس ہعورت گر ولی سے 
اجازت لے لفیرفسلم ےنا حکرتی ہا خی رفا ہراکرولی: کے مطا لق مرئنا نافذ نہ+وگاج بک ہنا ہرالردلیۃ کے مطابی فا 
بدجاۓگانگرد لکیئام بن کرانےکااخقیاد وکا لز الس ضصورت می اگ ری فا دفا شف ن ےی کیک وصالیٹڈکی سے ال 
کے و یک اجازت کے ایریا حکرلیا قمحا مضعقرہو جا ۓےگاالہتدد یکایز رلیرعدالت ییفکائ تن کرانے کا ار حاصل ہوگا۔ 
ال اش کے نز دک یا می سکفوکامفموں 
بے جا قا تک ایک وج کفو کے موم سے ا واققیت ہے بہت سے لوگ بت سارک چز 8090 
سے ھیں ج نکی یقرت نکلفات سے زیادائیں ہے دو کھت ھی کیم اپ لی کیا شیک طر نک بی ابھ تک یکول 
آئیڈ ہیل نی کالجنی الدا روہ بد اما نا نجوءز نرگی کے جملہو سک لف رھ ہوں۔ 
یش افراداس طرح کے تود سے عا جآ بیس اومجا رہ پور دارقرارد نے ھی اوردوخوداس بات ہے ڈائل ھی ں/ 
ا رح کا باج خودانئیں ن ےنیل دیاے۔اسزام می کفوکامطلب مال ددواتء جاوومنصب اورماد بی تکی بررکیکشیں ہے لہ 
اکر وافرادد نی !راغلی اخار سے برا ہی تو ویک دوسرے ک ےکفوی.۔(وساگل شہ ع٣‏ ال ۵۱۷) 
کفوژیاج بیس افنپارنسبکامیان ۱ 
اس ؛ وَاْرَبُ َعْصْھُمْ اكُنَءلِعْصچ وَالَصْلْ یہ قوْلْ عَليٰ الضَاَة وَالسَاام 
نول محمْیم فلس کلز کل : وَلَرَت رسیم اکس للا 
بقَببلة : وَالَوالی بَعْضهُمْ اکْفاءْلَعْضٍ رَجْل برغ رولَمِتتَر لفَاصُل یما 


جا کے 


من فُرَیشٍ لِعَا رتا وََنْ مُحَمّدٍ كَِلِكَ لا ان يَگوْم تَحَبًا مَشْهُوْرَا کَعْلِ بین 














فیوضات رضویه (طلاتم) 4۷ 


: لْجَلاقةء کاتۂ ان تَقإ للَااقة َتَسكبت لَلة .رو باھلةلِسراباْفَء 


عَاتة ارب ؛لَنَهُمْ تفْرُْقرَبِالْعَسَامَے ‏ 


چلرکفوہوت نب یس مت رہوگ کوک ا کی وجہ سآ لی ٹل ایک دوسرے کے سافن ےت کیا جا تا ہے۔ لی ق ریش ایک 
دوسرےکاکفوہوں گے ا ورکرب ایک دوصر ےک اکفوہوں گے۔ا پارے میس می اک رسکی ال علیہ کا بیفر مان فیادئ اگل 
ہے۔ ”قری ایک دسر ےکاکنو یں ایییلن دص ےشن سے ا دگرب ایک دصر کان ںای قلددصرے لہ 
ےتلتی ہے اود موالی ایک دوسرے کےکخو ہیں۔ای گآ دی دوصرےکاکخو ہے“ اس بارے یں دویا بی فحضیلت ممجرہیں ہوگی 
جوق ری کے درمیان پائ ای ہے۔ ا سک دش دی ہی وم وا نکر یں سان دس بیردای نول سے الوب 
مشپورہو جا ۓ یس خلفا کے ادا نکی خوانین ہیں( وممختلف ہوگا)۔ 

وپ ف 9ز کے عو و مک لد 
عربوں س ےکوی ہیں کیو و وکترہونے کے جوانے سے پور ہیں 

7ھ 
ب(١)‏ انصرجہ الحاکم بنحوہ عن عبدالله بن عمر۔'والبیھقی فی "السٹن الکیری' ۱۳٣/۷‏ والصغانی هو محمد ابن اسحاق کما فی ”بفیة 


الالسعی“۱۹۷/۳ وفیە راولم یسم عن ابن جریج وقد اخمرجه ابن عدی من طریق علی بن عروۃعن ابن جریج وعلی ضعیف حدا۔ وروی من 





ططرق کہا صُعیفة انظر ”نب الرایة“ ۱۹۷/۳ ۔۱۹۸ء ”الدرایة“ ٦٣/٦‏ 
ت ات کے اقتبا می خی اجما کا میان ۱ 
کافرمسلما نکاکفوڈیں ہو سنا ہتضوں نے کات تصرف دی نکااتھا وکا بھاہے او کی با تکیضرور تل مٹلاسیء 
ناف پٹھان جوسلمان ہودوسب ایک دوصرے کےکفو مین جمپورقلاء کے نذد یک( اسلام کے بعد ) مات ینب 
اورخانلدا نکائھلحاظہون چا کۓ ۔ حطر امام الوضیفہ دج ائشن کہا ےکی ریش لیک دوسرے ک ےکخو ہیں دوس رےعرب الن کے 
کفوڈئیس ہیں شاف اور حتف کےز دک کروی داش ہوں تذ خی رکفو بھی کاچ ہے کیک و بھی اگرناراس ہو فیا تن 
رتا کت 
سید ہکا ٹیرسید سے نیا کانفقبی مل 
علام ملا کال ین کا اتی ضف علیالرح کھت ؤں _یمعقد نکاح الحرہٴالعاقلة البالغة برضاتھا وان لم یعقد علیھا 
ونسی. بآ زابؿئل من با لغ ٹڑکی و کی اجازت کے بغیرش نیا حکر ےت زا ہوجاتا ہے ۔اخاف اور دنگ ارت ےکقوکاطٹبارگیا 


ہے ا کہ مت 












[ فیوضات رضویه (بل) 48٥۳(‏ تشریعات مدایے] 
ہے۔اہوں ن ےو را روم ا و ہا یغرم کہ اٹوم ام سار با پ ادا 
ے اجازت نہ نے ان عفرا تکوا رش کات ہے اورووقائشی کے پا یت شیا کا دگوئ یکر سیت ہیں اک زوا ہیس ہو تو 
اختاض ک۳ ک۔(داك سا:2 رو ہو ) 

اپ اورداد ای ابازت ہے رکفم نائ ناجائ ہو ای کےےقول سے اتیل سے سب کےمادیک پا دڑے۔ 
ق رن ید جش جن رشت ںکوترام قراردیامگیا ہے ال مل سید وکا خی رسید سے لاح نہ ہو نے کاوکڑیں ہےاددطاقی عد یٹ پگ 
یش ہے۔ مدکی رو گار ہو یں جلدری ای ححضرت علی ارم کا یک موجودہے۔ 

کیاف مات ہیں علائے دن ومفتیان شر تین ئل و یل می براوکرم جواب سےئع دلا لی کے مرف دم تازظر ایل 

() ایک ارت ہے بی دو ےا ےکیٹ نے جوا س یش ہے ا کیا نذا لکواو کک ف کت ہیں کاٹس 
کور ءکافرہواینی ؟1گریس بوانۃ کین والوں پرش ربج تکاک یحم ہے۴(۹) عورت الہ جوسبا سیدہ ہے اکر وہ اہ یامطاسی 
ٹس ے جونسا سینڑیں ہے نیا حکر ےر ائز ہوا انیل ؟(۳) ردیرسیر نے سیدوکورت سے نیا حکیا اور اگ روہ لکاح چا 
ہوا جواولا کراسل سے پیداہوگی وبا سیدکہلا ۓگ ای ل؟ بات ہروا : 

اماما ررض اش یب لوک علیہ الرح ہک ژں۔ ١‏ : 

لثواب(١)‏ حاشا را ےکف رس ےکیاعلاقہ ؛کاف یدالو ںکود بد اسلام با ےک بااوب مان کوکاف رسکی ہیں :امیر 
لن موٹ خ یکرم ادوچ نک )نے اپی صا اد جفرت ا کٹ مین پک حفرت بقل ز ہراریشی ایفدخنہا نیل امیر 
ال نین ع فار وق اض رشی اتکی عنہ کے اح یش دی اوران سے تحقرت ز ید ہل نعھمپیرا ہو ئے اورامیہ را سجن فا مادات 
ئےیں۔(٢)‏ سیدہ ا تہ با گر وک تی ےا ج سکفوے نا کر کی ہو جا ےگا اکر سید نہہوملا جا صد لق یافار وق یا ّ 
عخٹال ا علوی یا عباسی :ادراگر رکفو سے بے ا از ت ضر پجروٹی شا حکھر ےک فو نہ ہوگا تی ےکی شی انارک پیل ؛ پٹھان گر 
دہ مھزز ھا لم دین دہ (۳) جب پاپ سید ہواولا دسیونیش ہھنق وب مامت 

تنا مال بن یککھت ہیں۔ 

این اپنانسب چا یااورددس انب تاد باب لوم ہواتو کرات 1 سن ا یق 
نا حافصل سے اوراگرات کی ںککقونہ ہوڈاول اوت نیس ہے فور تکو ہے اوراگر ان سکاب ال سے بڑ کر ہے جو ایا یکو 
یں گور نے شو دواد اور انب دوس اتاپ ش ہکان لا یل ؛ چا ہےر کے باطلاق دید ے۔ اکر خی رکھو ےےکورت 
نے خود یاااں کے وٹی نے پا حکرو گر اس کا خی رکخوہونا معلوم تہتھا ا ورکغوہونا ال نے خلا ہرٹھی نکیا تھا تہ کاافیائیں کی 
مصودت می شور تکوش ودوس ری م٠‏ ا یکوئیس رکوزت مسجھسولة اسب ےکی غیرشریف نے نا کیا بعد می تر 
نے و یکیاکہ بی میرئیلڑکی ہے اود قپضی نے ا کی بئی ہو نے اعم دےد یا ا ری سکوائع لک رن ےکا افتیار ے۔ 





سور ا ےا 





فیوضات رضویه (جاتم) ۱ تشریحات هدایه 
(ماضشکی ری کاب الا) ۱ 

انام ھا شید کان می ہےکرقریش ایک ددسرے کے مل ےکفوہیں ما ور ب ایک دوسرے کے ل ےکفو میک رقریش سے 
لوس اسلام یس اگ یا کے دو ا پلشنیباپ داداءیا تن با پآ زادی شی ہوک رے ہو دو ایک دوس ے کےکقوہوں مگ 
مین عربوں ک ےکوی ہوں گے ۔شائی 

امام رض انی بر کی عل ال رح کھت یں 

سد ہق ہک حورت ےہا حکر سح ہیں ادرسدالٰ کا لاح قرلیش کے ہرقی سے ہ وکنا سے خواوعلوی ہو یاعباسی یا فی پا 
صد لق ا فاردقی ا عالی یا موی ہر نی رق ریش یی انار انل یا پان :ان یں جوعالم دجی مغ م سن بواس ے م طط اح 

:یکنا ہے درنہاگرسداٹی نبال ہے اوراس خی رق یی کے سساتھھ ا کا ا حکرنے ول وی پاپ یاداد ایس تو نا بل ہدگااگر چہ 

ایاگ بائ یکر ے؛اوراگر اپ داد اتی می ڑکیا ا ای ےئ پیہکر یگ ہیر اب ان کے ک بھی نہد گا او رگ بالقہ 
ہےادرا کاکوکی د ینیل تو دواپتی خی سےاس غیرق شف سے انا کا کسی ہےءاوراگ را ںکاکوگی دی کیا باپ داد رداداا نکی 
اولا ول ےگوئی مردسو جود ہے اوراس نے بش ازائ ام پش کوخ ری جا نکرصرا ےا ناج کی اجاذت دن دی ج گی 
ات ہوگاء ورنہ بال ٹکاکیا یا ہواگی اف لفحض ہیا انام سا اتل درقارد اتا یر تاب مع وذب اترک 
ری می تع دبجکر ہے( ف وی روگ ہکتاب النا) 

حافظط ای کیرش اض کھت ہیں - 

ت غزی یش ہے سو لڈپی٥لل‏ ال علیہ لف ر وت ا وت اک لرگ یک رسکوصلہ ری سے لوک تم ےعحبت 
کر ےنیس گیتہارے مال اورتہارئی ز نی می اللہ مرکت دےگا۔ بعد یث ال سفند ےر یب ہے بیرف مایاتصب نب القد 
کے ا ںی چلقا ہا فضیلت بت اور پرہیزگارکی ےق پ- 

: چ بخاریشریفاش ےروگ الد لی ول علیہ یلم سے در اخ تکیاگیاً اکب ےڑیادہزرگکون ے؟7 پ نے رای 
جوسب سے(یاد ہپ ہیزگارہولوگوں ےہا ہم بیعام با تی پوت ربا یالچھرسب سے بادوبز رگ نحضرت اوست علیہ السلام ہیں 
جوود بی تھ نمی ذادے تھ دادابھی می تھے پردادا نیل اہ تھے انہوں نٹ ےکہا ہم میٹجیئل پو تفر مایا قرب کے بارے 
می پو چجے ہو سد !ان کے جولوگ جاہلیت کے زمانے یس متاز تھے وی اب اسلام بھی بین یدہ ہیں جج بک د یکم دی نکی 
بے 6۔ص لکرلیں_ 

پا سکم شریف ہیس ہے ادق ہاگ صسودتں اور الو ںکویس د کا بگیتہارے ولوں اورکلو کو تا ہےمنداریش ہے 
حضوز٥لی‏ الف علیہ یلم نے ححضرت ابوذ ر ہےفر مایا خوال رک کسی سر دمیاہ رکوقی فضیل تل کت ہا تق کی یش بدوہ جا 

ْ فضیلت ہے ۔طبری یس ہےیمسلمان س بآ لیں ہی بھائی میس کسی رک فضیل تن کرت کےس تم سن بر میں سیت 


حا جو کے لے ات عو ہک ع اعت تح تک سے و یی جع مو کے ری .8ے 








[ فیرضات رضویه (جلٹم) 


سب اولادآ دم ہواورت وحفضرتآ یا سے پیدا گے گے میں لوکواپنے باپ دادوں کے نام پف رکرنے ے از بورت ا شال 


کےفز ویک ریت ک٤قدول‏ اور لی برندوں ےگھی زیادو گے ہو جا ؤ گے ۔ این ال حاتم یش ےتضولی ال علیہ یلم نے کہ 
والےدع! نی ٹوا سارہ وک طواذ افکیااورارکا نکوآ پ انی جچٹڑری ےجچو لت تھے پھر چون دی اس کے نٹھاےکوکہ 
زی قولوکوں ن ےآ پک اتھوں پا تھا جا راو رشن“ یل یی نے جاک رنٹھایا۔ انس کے بعد پان انی ای بوسوارہوکرلوگوںک 
خلہہ نایا نس می الل تھا ی کی پادکی مد دشا یا نم" کے نر ارگ شتول اوہ کےاسباب اور جا لیت کے پاپ 
دادویں ہن رک لن ےکیا کم اب دورکردیی ہے۔ 

ا وک 2ن نی ع2 میں ذئیلہ 
خوار ہیں بل رآ پ نے بی یت حلادت فرماگی ۔ جرف ایا ابق ہہ بات کت ہوں ادراشرتوأ سے اپے لے اورقہارے لے 
استفارکرج ہوں ۔ من راج بس ہ ےرتا ےنسب نامے دراص لکوتیککام رپ دا نی تم سب ئل برا سے ج رہ بت آیم 
سیلڑکے بس کسی فیا تی ہا فضیلت دی دنق کی سے ہے انا نکی برا فی ےک دہ رکیل :اوت ام ہو۔ 


و وماچتوھماجھسوو مور مویہ وو اش ٠‏ 


کن د یک دو ہیں چون سب سےزیادہپمیزگا رہوں- : 
: سندا یس ہ ےک جضورعلیالسلامتبر پر تےکر اییکینس نے سوا لکیا کہ یارسول اٹیل اش علی: لمسب سے یرکون ے 
؟پ نے فرمااجوسب سے(یادہمہمان داز سب سے ذیادہ یہی زگارسب سے زیادہ انی بات کا دبے ولا سب سےذیادہ 
برک بات سے دوک ے والاسب سے یاد ول یکر نے والا ہے۔ 
نچ میں ےتضودسلیاولعلیہ ول مکودیا اک یکوئی نز ماکو گیٹ بھی بعلائو سکتا تھا تھے وانے انان کےا ہیں 
جانا ادرتہار ےکا وں بھی خجردار ہے ہدایت کے لی جو ہیں یس رآوراست رکھا جا ہے اور جوا انیس دہ برا ہو 
ہے ہیں ۔ دوراب ال کی خیت ماف ہیں فضیلت ال کے اتد ہے نے اہ ننس پہ چاہے ہز دگی عطافراۓ یقام 
موراس ک یلم اود کیپ نی یں ۔ائ لآ بی تکر اوران احعاد رہش ریضہ سے استد لا لمکر کے علاءنےفربایا ہےک رکا ٹل 
ذیت ا رص نب شر یں سواۓ دن کے اورکوئی ش رط مت کی .دوس ون ےہار ےک ہ ہم ھی اورقو می ت کچھ ش رط ے اور 
ان کے انل ان کےسواادر میں جوکنب فی مرکو د ہیں او دہ میا نہیں تاب لا ظا می ذکرکر میں نلم داش 
ظفحت عبدالاشکع ے مردئی ہ ےک نول نے اٹم مم ہے ای لہ کو کے ہوئے سناک رٹ رسول انڈصی 
اویلےی لم سے بت اورتاملوگیں کے بہت ذیاد وقرجب ہوں لی فیا تی رےسوامی ل بھی بہت زیادوقریب ہوں النا ہے ہہ 


















۰ فیرضات رضویه (طلثم) (۳۵۷ 

موالی کےکفوڑیاج ہون اضف بیان ۱ 
اما الْعَوَالی فمَنْ گاج لہاان فی الاسلام تَصَاعِةا کون اکا یَبی لِمَنْ 
اه ؤیه .رن اَل يسَفی آَؤ لاب واج فی الاملام لا کون كُنْوا من لا 









1پ وَالجَة ء وائو بُزْمْق الَْق الوَاِجة 
اَسلم یلاکن تُفوَايِمَن لاب 
وٌاجنڈ فی الاشلام :را اشَفَحْرَِیْمَ بَ الْمَوالی بالاسلام َالْکَ'فَاۃ دُفی الْرَله 
تَطلرک فی امام فی ینیع َا فَگزت :لئ الرق اکر الکفر وفله تٹتی ال قِتتَرْ 
فِیْ حم اللہ 
تو ۱ 
جہاں کید املقی بے پٹ کے دویاپ شی باپاداد)لمان ہول ال سے زیادہ وں دواس کے ہپ 
ارہوں ےکن رخ کے جس کے پا ا داداسلام یس ر ہے ول اور شس پز ات خوزسامان ہوا یا ان یکا ایک اپ مان 
ہوالزیت دادامسارا نی ں )تو یف ا سکاکفڈئیں ہوگاجس کے باپ دادامسلمان ہوںں ینب باپ' داداکی وہ ےل 
بونا ہے۔ امام ابو یف ای ککودو کے سا تج شا کر تے ہیں جی اک تتریف مل ا نکا رہب ہے۔ جن بذ ات خودسلمان ہواہر 
وھاں کا نیس ہوسا جس کا اپ سلمان ہواتھا۔ ا لکیاوجہ یر ے : جھیوں کے ذرمیا انا لا مکی وج سے ایگ دو ے کے سائۓ 
تھرکاپپو ایا جا ا ہے۔آ زادہونے می بھ فو ہونا ان اورا کی مل د ونام و مت ہیں جواسلام کے اارے یں ہم ای سے 
پیل ذکرکر چے ہیں ال لک دجہیہ ہے :لام ہو ہجکفرکااڈ ہے اوراس می کت رہون ےکا مفووم پاباسا تا ناس بارے می ٤م‏ پهہ 
ہو کا اخقبارکیا جا ےگا 
شر 
محضرتعبدال یکن سعودف ماتے ہیں کین ایکنٹ نے ام ٹس نا کی ایک کور تکدنا کا پا دیا۔ ام قیس نے بیشرط 
گی کرت می اجثر کر کے لوق تم ےکا کرلو ںگی۔اتہوں نے بجر تکی اوران دنو ںکا ام ہدگیا۔انکو لوک مہاجرام 
تی سکتت تے۔(طرا یہی 
اکی پرعلا سان تھرنے اعت ا رما کیج قیاس ہے۔ اس داقہکوسبب ارشاٗشبرانا درستٗنشل ال ۔ل کردا ثوت 
ضمردرکی ہے۔اورردایت سے ان اگوی شجو ینیل _ 
ای ط رع ان بطالیمشہورمحرث نے متوالہاین ران می بتاک اسلام سے یه ع بابلا کیو ںکا نیا یل کےلوگوں 





ماب 








فیں ضات رضویه (جلٹم) 
یکرت تھے ےت نت 7 اوروں ے 
ہوجاۓے ۔ ا پہ یرارشادفرمیا۔ا روگ امیا جا لگاگیا د کرای و ے پپایٹار را یا یکنا کرانلو نے الگا 
روایت پپاظلائ پالم اسے سیھب راا۔ مہ جواب ہی وی کھی پل کت ہ ےکر جن لوکویں نے دہ جتیس کے داق وہب 
ھپ را یئ س پھیکوئی روا یت مع تی ہوگی- 

علام لا ڈال من شی علیہال رح کھت ہژں- 

جوفودسلمان ہوالچنی انس کے باپ+دادامسکران نت دوا کافس ج سکاباپ ران ہواورج٘م کا رف باپ سلمان 
ہوا کاکنڈیس جم سککادادایھی مسلمان ہواور پاپ دادادوپشت ے اسلام و وق اب دو ری رف اکر چرزیاد پچ سے اسلام ۶ 
کفوہںگ راپ دادا کے اسلا کا ابا رٹی رب میں ہ بعر لی کے نے خوضسلران ہوا اپ ٠‏ داداے اسلام چلاآ تاہوسب برا 
ہیں۔ادرم رت اگراسلام لا یا قد وا مسلما نکاکخو ہے جوم رت نہہداتھا۔( درا ہکتاب الگا ) 

امام اضرضا اتل بر یلوی علی ال رح کھت یں 

الہ یرکن و کےلعی شرمام ہی سک نہب یانب با پیش با چپال لن ہش ایی اک ہوکراگ سات دا لکا کا اگ اولیا رکیل 
وی اع تک دعارہو ںیھ جال خیالا ت پربی ئوام یں دستور ہےک فا اپے بر کواچا نویک ہیں + دوس توم 
دان وا اگ چان ےکی بات میک دہوفیرکن کھت یا کاش الا ناہش ی شا صلی ہد رد تی کواپناکفوضہ جانے یسید 
بواد وش صنر لق بافاردقی ماق ری کناچا گنو تھے عالائکحدبیٹ مل ہے۔قسریسش بسعضهم اکفاء بعض مض لیران 
کے ےکفوہیں.( فا وکی رضسو یی ےکتاب الا 
دی داری یںگقوہوتا 

قَالَ طرَنْعبَرْلبَسافی الائی4 آیٰ اليِیَانَةء وَضْذًا قَوْلَ ابی عَیيْقة وَآِی يوْمُتَ 

رَحَمَهمًا اللَهُهُوَالصّسِیْخُ ؛لَنه ین آغلی العقَاخِرِ ء وَلْمَرانعَْربفِسْقِ الزَرْج لوْق 

٠ نے‎ 


مَا نَعیْريضَعَاَتَتيهِ وقال محمد لائْمز :1ن ین ار لاجر فلات عَلَيْه 
اکم بن بل رڈ عو بضع ریز رج لی وق کزان ریب یو 








گر وی 


الیْبَْانُ ؛ ؛لنَه مُنْعَعَفٌ یہ : 
تم 
مصضفڈاتے ہیں :اس پارے میں دی نکابھی اطتبارکیا جا ]شی دجدار ہدن ےکا" 7 02۳080 
ے ےاوریی بات درت ہے کیب ے بدئیقاط رز اورکل ود تکارش برک وھ ے عاجسوں 









فیں ضات رضویه مِ۸ث) 4٥۸(‏ تشریحات مدایه ( 
کر ےکی ا سےزیادہ نی عار وو رن بک وہ سو یکر ےگا خجفرباتے ہیں نیہ پچزممترکی ہوگا یک ایک 
۱ تمکی؟ خرت کے امودسے بت دیائ امام اس پٹفییس ہوں گے_٢‏ ماگردوکوئی ایا اس ہو عماج مارے جاتے 
ہولای ا کا خراق ایا جا تام یااسے بازارکیطرف نکی حالت مس لا گیا ہیدہ بچوں کے ساتمدکھیاناہو(ۃ مھ ختلف برا ) 
کیوککہ اس کےتقجر ہن ےکی دلیل ہے۔ ۱ ۱ 
امش دیدار کات پیاادیۓےکایان .. 
ریت یرہ شی اللر من یکرمسلی ال علیہ یلم سے ردای تکرت ہی ںک یآ پل ان علیہ یلم نے ف رمیا زعورت سے 
اجب سے گا کیا جات ہے؛ ا کے مال کے لئ اس کےتسب ونسب+ اس کے جمال وخولصورلی کے لے اودد نی کے 
لئے ۔ لہس قودین دا( سےا کر کے ) کامیالی حا کر تیرے ‏ تح فا کآلودہوں .2س لک ہکتاب اللاح) 
عفر کول من سعدباعدیی نے با کیک ایک صاحب( جو ال دار تھے ) رسول انیل الہ علیہ یلم کے سان سے 
گزررے .تفر مل الہ لم نے اپے پا موجو اہ سے پوچھاکہ کید اشأٹل ہے؟ محابرنے عو کنا کہ ریا لان 
ہ ےک راک میفکاں کاپ مکیچجاذ ای سے نیاں اکا جاے :ا کیاسفا لک تقو لک سفار قو لیا جاۓے :اکرکئی بات کے 
زور ےک جاے ۔الینے یا نکیا ورام ال علیہ یکم ال پر چپ ہورہے۔ بج راک دوسرے صاحببگزرے,جھ 
مصلانوں ک فرب او رتا وگول می شا ر٤‏ جات تھے ۔آ تحضر تلالد علیہ ریلم نے ددیا تفر با اراس سییتخاق تہار 
کیا خیالی ہے؟؟ معا نے لک یاکہی ال ئن ہک اگ کے یہال اپ کاپام یتال ے ثکائ ندکیا جاۓ اگ کی 
فا کر ے2 ای سفا ہش قبول نکیا جائے ؛اکرکئی بات کت اگ بات نہک جاے ۔آ پیلی ال علی نے ای پفرایاءے 
ٹس ایل پپلشٹ کی لح دنیائرے بہت ہے ۔(یفارل) 
معلوم ہواک کو یس درائل دینداری ہوا ضرورکی ہے ہکوئی بے دی نآ و یکنٹاتی بذامادار ہو ایک دیندارگورت اکنوِں 
کنا بیع مردوں کے لئے ہے بہت ون ےکا مطلب کہ ال مالمدا کی ط رح اگرد یا نج رکےلوگ فر کے ج ایق ان سب ۰ 
۱ سے براکیلاخر یٹس درج یں ہوم ہے در عد یٹ شی ںآ یا ےک رجب دیندارلیگ مالداروں سے پا سو بریں پیل 
جن ئیں جانمیں سے ر 
علا ان ھا بن شا ٹ شف عل ال رح کت یں _ 
تھی عامجا ل۶ کو ہوا کی یی شرافت اقوی وارنع ہے :اد یوں ہی عالنقہوقدہ جا لف اک گا او ہیں ی 
یترٹی عالم جا علوکی اود ال ترٹیکاکخو بنےگا 
لق رادرنپردی رحاش جائع الا ما قاضی خان ےمقولی ہنی عا ا مر اواب لو یکن ےکک یھی 
شا اہی پرغالب ہے :اود دش ہ کبزا نے اس برجم کیا ے اکا وی رونے ا کوپندق اہ اورا سک 


ول 








ربظاہرے۔ 
سط میس ہ ےک ھا ہعلوی لی کاکنو ہےکیونگجہدہکی شرات اتکی ہے ار اورفربا ری نے مریدذکرکیا یط٠‏ 
زی فی جائع اوک اوردرنے ا پ جن ممکیاہےء 
اور فساوی خیسریے لنفع البریه ےکقرت ای ع اس ری اث تھا مان فر مایا ِعلا رگوعا مم ون برسات< 
ورجات/2 گی اد ردودرجول ‏ پا سوسال یکا سر ےادداس پراماع ہے اورتا مھ کنب بی ھا کم کے نمس 2 
س :چینشقواکی نے اپ ارشاد کیا عال راد چائل برا ہیں م ترٹی دورخیرقرش یکو تفر انی فرالی- 
۱ : (رتا تاب الفاع) 
ال کے اخقپار کو ہو نے ےکا میان 
ال 5پ تر ہفی الال وَمرَ ان بَکڑم مركا لِلمھْر وَالَقَة وَهٰذا و الْمْيَر 
فی گاھر الرِرَاَةء عنی إَِ من لا بَِْكھُمَ زا يَمْيِكُاََتحُمَا لا يَکوْْ كُُوَا 3ن 
مھ کن الع 0ڈ ین رنقدہ رَيالكَدفوَامُ لازدوَ ج رَففۂ .رَالْمراهيالمْر 
کڈ کا تکارَُرا تَْحیلۂ :َو ما وَرَاءه مُزَجُل عرْكً .وع ابی بُمُق اله اعْتبرَالفُذرَۃ 
غَئی النَفَقَة دز الَْفر ؛نَه تَجْرٍی الْمْسَاعَلَة فی المهُر وَبعَد المرْء اڑا عَلِْ 
يسَاراِنه ۔ ۱ 
رہم 5 : 
٦‏ ای می ھی (کخوہہونے )کا اغتبا رکیا جا ۓگا'اوراس سےمراد یر ے: ویشفس مہراورخر کا اداش کاما نک ب۔ اہر 
روابیت کے مطا ای ری باتہم مجر ہے :ئا کک ہج ان دوفو کاب اک تہب یاا ان دوڈوں مل ےی ایک کا مالک نظ 
ووکفوئیں ہگ کیڑک م رضخ کا پرل ہے ںی دای ضروری ہے اورخر کے ذ ری ےکاروہارحیات 2 ہےاور رتراررہتا 
ہے۔ہہرے مرادددمقدرار ہے بوعا م ردان کے مطابی لی ادا اتی ہے کیوکہراسل سے زیادہ ہو ہوگادوعام ردایت کے 
اب سے مو ئل ہوگاامام داسف سے ببردا تممقول ہے :انوں نے صر خر کی ادا گی پقادرہدن ےکا ا مارکا ہے ہم 
کا انپا سکیا کوک یش سبولت فراہ کن کا ردان رگا ہیام ردکا اپ صا حب حیقیت موق مروکہ برک اداشگی پرقادرشار 
کیاجاناے۔ 





فیوضات رضویه (ممم) +٢٢٢(‏ یھ 

بای دیشر کےکٹوہونے می پشی جات 
علاساکن ابد بن شا شیع الر کھت ہیں۔ جنلوگوں کے پ ذلیل بے جاتے ہوں دواٗھے پشردالوں ک ےکوی , 
لا جرتہانے دالنےہ پا پچانے وانے. ساس ہچ واسے بیان ک ےکوی جکپٹرا یت طرفرش کرتے اتھادم کرت ہیں اور 
اگ رخودجوتانہہناتا ہو کا خاش داد ےکا کے یہا ںلو گنک ہیں سیکا مکرتے ہیں یادکاندار ہ ےکر بن کوئے جو تے اور 
بات تج وی ر+کاکخو ہے لونہی اورک موں میں ۔ نا جات زنکمو ںکی نوک کر نے وانلے پاوو وک یاں ششن میس الکو ںکااجاح 
کرنا ہوتا ےہ اکر چہر رسب پیٹوں سے رڈیل پیش ہے اودعلاۓ عق جن نے اس بارو ٹس می فی دیا ھک کہ چہ کے ی 
ادا ہوں :اج وظی رہ ےکوی مرو فا مر تکامدارگرف دخوکی پر ہے اودائی ز مان شک ددیاخت پیلزتکامد ای بل 
اب تزد نوک وجاہت جشکھی اتی سے اود یلوگ چوک یرف مل وجاہت دالے کیچ جاتے ہیں لاملا متاخ بن نے ان کےکفو ٠‏ 
ہدنےکافکی دیاج بکرا نک نوک یاںعرف می ذ یل نہوں۔ اوقا فک نکر یبھی جملہ پیڑ کے ہے؛اگ رز لکام ردق 
ج ہی نوہ وکنا ہے انی عم دبین پڑھانے وانےت جروخی رہ ےکفوہیںء بھی فضیلت تام اتل پرغااب ہ ےکنا 
دی روھال کےکفڈئیس.(رفتارکتاب الکاع) “ 
فا تکابرارعرف دتیویی ہرے :اعد فی 

فا ء تکا مرا رگرف د نوک ہہ ے۔ ال اعد وکی دضاخت یی ےکفوہونے یس جقت بھی انقبار کے جاتے ہیں ہش ن اتل دیا 
سے ہن ط رع مالی پیش ارت کے دمکر را نو ان قام دتیاوکی شعبہ جات مس دخیاوئی عر فکاانقبارکیا جا ۓےگا۔کرال 
اکس شع کو چ٤‏ د پت ہیں اور شع تق رجا نے ہیں ۔لہذ الام کے اجکام ش مرف دنیا کے ابا ےکفوکااقبارکیاجاے ٠‏ 
گا ا ورای قاعرے کے مطا بی دنیاوی شع جات تحاق یکئی جز یا تکاانطبا قکیاجا ۓگا- ۰ 
ونٹھالی کے اتتبار کغوہو ن ےکا ان 

مان الْكفَاء فی ایی مر ِیٰ قزلِ ٍى عَِقَةوَنعَمي رَحمهُمَ الله عَی ِمٌ 

موق فی الیسار لا بُگاُِها القاوز علی المھُروَالكقٍَ رالاس رون بالیٹی 


سر و 


ا ای تھے سی ۶ہ کی ا و وی کا کا یب ھا و 
وََتعيرُوْنَ بالْفَقر .وگال ابو يُوْسمُتَ إلا يَعبَرْ ؛رلنة لا بات لَه إِذ العَال عَاج وَرََخُ 





بھی 
بہرحالی ہا ں کک صاخب حیقیت ہونے کے جوا نے ےکف تلق ہے امام وعیفہادراما مد کول کے مطاقن ا کا 
اختارکیا جا ےگا۔ بیہا ںک فکہرایک ماندارکورتکاکنو”ش یں ہوگاوصرف مبراو مھ ہکی اداشگی راد ہوا کی وج ے.دہ 
صاحب حفیت ہون کو گکننوکی وج خیا لکر تے ہیں اورافلاس اورشر قمکوش من دک ی گت ہیں ۔امام ابونیسف فرماتے ہیں نی 


٠ 7‏ ٹر 








[ فی ضات رضویه (مِلانم) 
ْ ۱ پارے میں صاحب ضیقیت ہونےکااننپارکل ہو کیونکہ ا ےےکوئی شبا نیس ہے کیوکمہ مال نے جانے دی یز ہے- 
مز تال غغل۷ذیىخ+م ۱ 
ْ علاءعلا الد یئ اتی علیہ الرح کھت یں ۔ مال یش لکغاءت کے عق ہی ںکیی رد کے اس اتقامال ہدک ل اورنقتقویۓۓ 
قادرہو۔اگر پش ت/تا ہو ایک نا وکا فقتردیۓ برا ادربوہورشہرروزکی مرددرگی انی ہوکگورت کے روز کے ضروریی مصارف روز 
رے کے۔ ا کی ضردد تما لک مالی یا ہیاس کے برابرہو- 5 
رد کے پان مال گر تنا مہر ہے اتفا بی ا پرقرخ بھی ہے اور مال اتا ےکی تر اداکردسے یا عن عبت کو ہے۔ 
عور تنا ہے اوراس کے پاپ ہ دادائھی ایی بی ہیں تو ا کا نکی بششیت مال ددی ہوگاک ہہ ٹل ادرنفقہ دتے پقادەد- 
ماندان کا نابانغ ڑکا اگ چروہخودما لکاما لکن گر ملندارقر اردیاجا ےگ کچھ نے ہچ ءباپ:دادا گول سٹک نک بلاتے 
میں جختا نے کا حکیاادرقدرت نے مبرمتا فکرد بات وکفوئیس ہوجا ۓےگا رفا رت اتا رشب خقد او کے تہ 
کفون تھا ۔افقہ برندرت کو ہونے میں اس وقت ضرورکی ہ ےک کور ت تال جماح ہوہ درنہ ج بکک اس قائل ندہوشھ ہر برا لکا 
نتر واج بی ؛لپذاس برق رر تک ضردری یں صرف رٹل بھ مت ۷ل ے۔(مت کاب لا) . 
علا مان عا بب شائی شی علیہ ال رح کھت ہیں۔ : 
پ نے متلو مکریا کیب ددائل مر فکاتقیراننا اذ ای بات پ داد ہوگااس لئ اگرکوئی امی حا باا کا ناب اور 
مالداراور یرہ ہواورلوگوں جل رپ وال وو کٹ ینوی :یٹ ےثورت ماخسو فی ںکرق جیماکو+دپار]ًارولاے 
وغیرہ سے جاسؤ ںکرثی ےاگر چرھاکم اودا کا نام لم کےطود بر لوکوں کے ما لکھاتے ہوں یہ یہاں دار اگ ظا رد 
رفعت سے۔(رفار باب الکفاءۃ داراحیاءالتر اث العربردت )٣۳۲۴۲۴‏ 
ےک اقبار گنو ہونےکایان 
(ه نُعْتَر طفی لكَتاع) وَهذَاعِنْة ای مُت کم رَحِمَهُمَا الله .ون ابی 
عَیبْفَةفِیْ ذِِكَ رِوَایتان وَعَنْ ابی يُوْمْفَ الا تُعبَرإلَ ا تَتْحْش تَالْعَجّام 
َالْعَاِك وَالدبَاغ وَجْۂ الغتَارِ اق المَاسَ َتفَاحَرُوْم بِحَرَفِ الْجحرَفِ وَبَعَیرُوْنَ 
ِبِدَنَاءَيِهَا رخ اَل ار اه ة لٹ پلاوتؤ. تنک الع نْ 
الْحَيسَة لی الْقَيسَة مِنه 

رم 

وو کا بھی انبا کیا جا ۓےگا امام ابو بییسف اوراا مگ کے ندرک ہے ۔ تی اما مابوضیفہ سے دوروای تنقول 


سیے۔۔_-۳ 


فیوضات رضویه (بلش) ۲ 
یں سا ماما وبیسف سے پروی تھی منقول ہے :ا کا انتبارصرف ای صورت ش لکیا جا ۓےگاجب مرداسے پیٹ اتارک ۔ 
تےکر ھا جاتا ۂ جس ےنا جا ےکی دباخ تکرناو یرہ لکومعت رک کی وہہ ہے :لک پیٹ کےا 7 
حاے گی بھی طدد پولیک دوسرے پا رکرتے ہیں اود پیک ےکترہون ےک ہج سے ایک ددسرے سے عارخسو ںکرے 
یں مادص ے تو لکی تچہیے ے: یت ات رپے دلی زی اےتید یکر ےکا کے مقابلہٹ کوک اچ پٹ 
افقیاریایا٣كاے-‏ ۰ 
لاہن عابد بن شی تق علی ارح کت ہں_ ۱ 
جن لوکوں کے پل بے جاتے ہیں دو اھ پیٹ والوں ےکوی ہوسکتے ملا جقتابنانے وانے( مو چی) پل 
پچانے والے اش چود اہی مزاطرفر وی ویر تا جروں کے اج ن کا پیش دناوک انقار سے شرف چیڑ بنا جا ہے ۔کفرآیں 
ہگن ۔(رفتار کاب اللکاع) : 
ا اح دضاتقی ‏ یی علیہ الرج کت یں۔ 
لاک ہوتے ہو ئے ما لاگ ریم بالغکا کا ںکقیمیہ سے ان تن ےےکردے یا اما دخ ازن7ایاطارےرےڑؤں 
ا 5مافندلائم ہےہ پچ ا ھائی وا اعتران فیس جیا فو ےکیا ہو ٹس خرہب بانسب یا پا للہا 
پیٹ یس ایی اک یں جس کے ساتھداس دن رکا کا ان کے ول کے لئے با عح تک وعارہبدنا نی ہو اگ ریا از یا برگا ول 
ورگ یہن بالفہ مک تیم دق ہول چا اکا نے خی نو بی کے ایا کردا ہوائ یں او رکفو ےار چا 
در جودل قرب ہوا لا اجاز تپ لف :ےگا رہ/دےگاردہجا ۓگ جالزآرد ےگ پائڑے_ 
اض کاہرؤئ) 
جب با خودا ںکرن جال کوکورت ےکرک ہ ےیور تک جانب سے اک عصورت شی فا رت معت ریس ۔ چتن 
قرت دا زی شی التلل خنرنے ش یلو سے جو ری ہا دشاواما نکی لی یں ماد کی اور خر تم فاروق نشم رت 
تل عن کے ہدیٹل اییان لی ادرنبا نس دوفو طرف ےکنوہونےکانقبارہے۔ ۰ 
جبکورت یشک ےکم رکےیئوش میں شاو یکر نے نر 
َال و ََحَۓ لَمر رٹ عغ مر لھا زا خیزام عیی بن 
أِیْعَقة عَٰىييم ا مََر یه ربکا ھا4 ولا کس لم دک ََعة رمع 
متخ لی گل مُعَمو علی اغتار قزلہ الْمَرْمُُع ال فی النگاج یر ان . 





۹ می جوا 





کے 


. 
زرسادرغی ۵ق _ _ جس  _‏ تشریحاتدمات) 
ٴ 


وڈ صَحّ ذِكَ وَهلذدہ شَهَاَةً صَاوقة لہ .هک ا تا وا لی اْعَشَرَة عَقَھا رَتنْ 
آشقَط عَقَہلا حرط علیہ كَمَا تد امم وََبیٰ عَييقَة ا الَزیاۃ بْععرزَْ 
او المَھُر وََتَعيرُوْمَ بْقصَايہ اب الْکفَانَة پخلاف برا بَفة اللَسِيَة ؛لَنَهلا 





2.7 
تم 
فر مایا :اوج بکوئی عورت خودشاد یکرے اور اپنے ہریشل سک مہ مقر کر ےق امام ابوحفیفہ کے ند یک ایا کے 
میسو ںکواس پراعتزائل نے کاقی حا +وگاج بتک دومردا عو تکوموشل ادا کرد ابا ال ورت سے مگ 
افقیازکا لک رلیتا۔امام او یسف اورایا گر ہیف بات ہیں :ایس اس با تکااخیازکیس ہوگا۔ادربیگی امام ٹہ کےا قوگی کےانتبار 
ےک ہوگی جب ا کو ا سقول پرانقیارکیا جائے'ج٘ سک طرف انہوں نے دجو غحکرلیا اک روٹی کے یناب ہوسکماے اور 
بات درس ئگ ےےاود یبال بات ہم گیا ہے۔الن دوفو جحقرا تکی دی ىہ ہے : وس ددم سے ابی ژائرہوٗووال 
عورت کات ہاور جیٹس خودا نا قکوچوڈ رے اس پاعترض فی سکیا پاسکتاجی کہ مق رک نے کے بعد لاے ماف ام 
کیا چاسکنا ) ہے۔امامابوعطیفہکی دل ہہ ہے: نحورت کےہ رپس ت ہر کےزیادہ ہو ےکوقائ تر کے ہیں اوراس ک ےک بہونے 23 
' وارسؤ ںکرتے ہیں تق ریگ گکف کے متابہہ+٭ جائۓےگا جہاں کک ہہ رۓےکرنے کے بعدمجا فکرد ےعلق ہق اس بارے 
ماس ںی کی جانی۔ 
ش‌ 
امج رضانٹی ب لوک عل ال حم کھت یں۔ 
الہ پرولا یت ہر بی یکویس ہو کا ہرصب ےنتف فیک یادد کے دادابردا کے اولا دش جومردعائل با ہورشے پے 
می کا ہوا سو لا لاعورت کے پرداداکےسو تی پردادا کل یں پت ےکاپچتاء جبکگ الن ئل ےکوگ نس ول با 
موجودہ ما ںکواصلا ولا یی +اور بعد بورغ ا ںکوولایت ےکو ۰ات بل خوا وص سوجودہو ینوہ 
' (نارق ضر يتابالان) 
علا اہن عاب بن شا نعل ال رح مھت ہیں۔ 
اس کے بداو کات احتر اض صرف اس صورت می سے جب لڑکی نے فی رکفواوراخچا یک رئیا کیا مو یاجب کا 
ےڈ و یکو خی رکٹ ہونےپاعلم ہوا نة صراصث اس نے اپقی عد رضا کا انہارکردیا ہو ا کا فیا پاش لک رن ےکا ہے اورقق 
اھت را بھی صرف اولیا ءخصيوحاضل ے سی دسر ےکوی ء(را رہاب النکا ں 





سے مم 





مَھر امْرَآیہِ 





الَْفْة مِنْتَمتا ؛ هو الرِلَامَة يك بيِفَرط اکر نک فَرنہ يك التلة ء رَعدَركَه 


رج : 
جب اب ان نان ٹیک گا کرد ےاوداس کے ہہ رخ شک کرد ےا اپ ناباغ کا میا عکروائے اود ا لکی ہیی 
کےہ ریش اضافرکردے ان دوتوں کےقی یہ بات جائذہے۔ با پ یاداداکےعلاوہواو دی کے می ہہ بات جانونڑیں ے 
امام ابوحفیفہ ک دک ہے ۔صاتلن :یف رماتے ہیں :یرگ اودذیادئی جائز نٹ ماسداۓ اس صورت کے مل یکی یش کا 
خسار ولگ برداش تک لیت ہیں ۔ ا کل مکامف بد ہے ہے :صا این : کے نز دسیک دو منقدسرے سے چا ناس ہوگا' کیونل ولا یت 
میں شفقت ضروری ے اورشفق تکی عم جد یک وجرےعقد باٹل ہو جا ےگا“ اوري ای لے ہےکیٹرنل سک ےگ یکر ن ےکا ً 
حفقت ے رؤحلزنیں ہے لی اکہسودے یل ایا ہوتا ہے می وجہ ہے : پاپ اوردادا کے علادہ اورکوگی اس باقن کا ما ہیں 
جھتا۔امام ایی لی مل بے گم۷ ماشفتتکی دییل پر ہوگا اورووق ری رحۓ رارہونا ہے اور کا یل یہ مقاصدہرے 
بپڑک رہد تے ہیں جہاںکک ال ےۓتعل ق ‏ نے پتتطن ہے نذووصرف بای تصرف می نقصددہوتا ہے اور( شش تکی ) ول (لتن 
تر ہچ رت دادگا) ہم نے با پ' داداکےعلاو دی محددم پائی(قزاس وج سے ان دووں کے علا دو یش دی گ 

شر : 

عم ابع عابد بن شا نی تی علیہ ارح کھت یژں- 

اگرڑی نے خودی خس سے لڑ' بھی فا کرل ا میں معلوم ہواک ہو ظلام ہن لک یکوخوداختیارن ہوگا انس کےاولیام 
کقی نج ہا ادراگراولیاء نے تودٹیا کیا کی رضامندی سے اوراولیاء ن ےکفا ہتشر ےکک با کا کے وبت ز وج نے وتت 
سے 


و ...سک 

















زیوضات رضویه (جلاگم) ج۲۷۵ تشریعات عدايه 
اح وا کوک ون ےکاخ دک اک شرطپاولا نے ا کرد بعد مل ےکا خیرکفوہو: نا وا تذاواا رکون کااناہدگا٠‏ 
نا ہر ےکہ یکحت گار ادرشموت اترام پٹ سے اورظا رکیے نہ ہو بی زاریش رستلیمصوط ےعقول جن جو خی 
سے ےت رقرادد نی ہے اک یہ نا ٤ۃ‏ لجا پجبا لزا شا ۱ 

اہن انی علیہا حم کھت یں۔ 

نے جب خر یددفروخت یا نا غکر لات یا مودو لکیااجازت ہقرف ہوں گے ماوراگراس دی نے چ کے و سے ۰ 
خی ؛ازت نر دگ ولک اپ جو کے بعدان ام نفک رکا ےکک قوف تاس لے صرفلڑکے کے مو سے 
نز ہوں گے اوشقرا ایال مار ہے پاکرہ پل اگر اپ اع اعم نے بر اٹل رت کان بل 
بوجاتاے اود بضرپجاس میں ہوااک شس کے اخ نک بای ضر ےگا اکر چردوال مناٹی جائل ہو- 

ال تہات) 
ہر کی یازیاد رن میں امام صاحب واج نکاخلاف 
یں معنف نے بی صنلممیا نکیا :اک کوک باپ اب با لکائا عکرا ےاوزا کا مرکاکرتاہے یلا بائن ےکا 
یں کرت ہو ا کا مہ رز ید کرد ادف شی جئ ہگ یکن پاپ اوردادا کے علادد ای اکر انی دوسرے 
کے لئے جا نزیس ہوگااور لیذ کے ناد یک سے ان :نے ہہ بات :یا نکی سے :دو ود ہرک منقدارش 
کی انال مگ ہوکنا ہے نا لقصان لیگ عا طور بر داش تک لے یں .اس حا تکاموئی مب ہے ہے صامجی نے 
زد یک ایاعظد جا یں ہوگا الیاجیے: :پاپ ادرداداار فکار کی ای لے دی گیا کال مل أپقاز یئ یق اپے 
لن بچوں کے لج شفقت فقت پالی ای ہو۔اور ہا :ان ددفولنصورقوں مشفقت شذق تکامپوممنیس پاب جا ال جب شخقت معدومھ 
جا ےگ کے تج می عق تر اردیاجاۓگا۔ 

امام لولینہنے ایی دا جھ رکا راز شفق تکی دم یل پوثااوریق بی زی ہونا ےشکا یس بی قاصد ہدتے 
پیم ظا ریا قن رت ہاج شیرف وخت م تر فکرصودت اس ےتلف ہد ہے 
اپ :لن یا ےگ شاک خ سے 

فوَمَنْ رز 32 ابْعَأرَھی صَفْرَة ة با از روج ان وم صَة 
سا4 :لن الاعْرَاض عَنْ الْکفَاءَةٍ لِمَصْلعَة 


تر رَمنتمت مُرَصَرَز مار آقدم الكَفا2 لاجر . 








سی الله عَنه هوَهْذَا عِنْد ایی 











7 


[ فیرضات رضویه (طلٌ) (4۷۲۷ تشریحات مدایاے) 


شی ای بی جونا نم گی شادی می لام کےساتموکرد ےی اپنے ےجو نبا کی شاد کیرک کرد ےا 
سے بات جائز ہے ملا ما لیف کے ز دی بھی میم ے ا لک وعہی ے :کٹوے اع رن کر اسیا ای صلح تک دجرے ہوا 
جوکئو لئے مات نز دیک ی فا ےج ظا ہر کوکہیہا ںکنریس پایاجا تال لیے بی جائڑیل ہوگا۔ 
یکا فس٤‏ نہد جآ زادکیاگ یا7 واصلی اد ہے اور کا با پآ زادکیاگیاء ور 
اںکا گ2 یں اب سکادادا 1 زاریاگیااور: نس کادادا؟ زادکیاگیاووا کا ُکنوے' کی زار یت سے ہے۔ 
بی لونھکی کے آ زا دکرنے وائے اشراف ہہوںہ ا ںکاکخھوویں جس کےآ زادکر نے والے ٹیراشرافی 
ہوں فا یھ لیک لاو کر چرداڑک خ شقن ہد۔اواہ رن اعتقای ض کے بدد جہابرت اڑا 
٥نی‏ کور تک اکفودوبد نرہ بجی ہکن جم سک بد خابی ح رکفرک نکی ہوادرج برمروب اپیے ہی کا کیب مرا یک نی 
ان ےت ماع یی ہوک ناکود سلمان بیس ہکٹوہونا گی بات ہے چی ردان دوہ ذ ما ہکان کے مقائکز 
اقوالکابیان حص ال یش ہو چاہے۔(عال میک نتحر ف تاب الا ) 
یی نے ابی ببل ولرک نے گان کیا لڑکاصان رای ریس ہدش اے 
۴ شراب کا وا وگ پا یاد یٹ ا ہگ ہوا ریگ کم ا ماپ راشواہیں ہیں اک نصورت می گر با پکا فا 
کے وقت شر لی ہدنام روف نہ ہواور ا لککاغا اب خاندان صا ھن لوک ہوں و نا ا ال ہوک ین ای وکنا اورے 
منیلہ تفقہ ہے جیا کروی ےاہتاماورما مین کا لاف ا صورتائمل ہے جب گا کے رت ا پک 
لڑ ےک رکفو معلوم ہوم غیۂ شی اتکی عندکےنز دک یا ا ہے وک با پکا ھی ہے اویل 
صاحبالراۓ لہ ااکرنے انچائی سورد بچارکیا لا اکہیرفیرکنوکفودالوں ے؟بتر ہے ہج ٹ ایی ےی ے۔ 
(تار سے الباب الخامس فی الکفاء ة را کب نادپاور) 
اہر کن اعتقادی 2بد دردی) ئن لے داد اپ رود دیز نل 
بی کی بدڈی حدکفرنک نکی ہداد جب ذہب ا ہی کا نک بدڈائی عدکف ککپیہوان ت ریا ہو فی کا 


کو سان یئ کو ہوناتھ کی بات ہے۔یے روہ *د لی زمانہکہالن کے عقادواقوالی نے یس اسلائیبرادری ٹل 
ر نے کےےقائل می ضرکھا۔ 


7 سمش المشرکت حمٰی یومن (البقرہ (221 
7 اورک دا یورتول سے کا نکر وج بک سان د+وچا میں اور ےئیک سلران لو“ اش رکےاھی ہے۔اگر چہ 


سے _- ہد 


: 


990 









[ فیرضات رضویه (طك) 
و یں ال بواو را دو کاشروں کے کا شش مردوج بتک دآیمان نہ میں اور بے شک مسلمان خلا م شک سے اچ 
ہے اکر چد ہیں بھا تا و دووو زا رف بلاتے ہیں اورالل جن او مشش کی طرف بلاج ہے ؛اپےعم سے اورا پت یآ جتیل 

َ لوگو ںکییے ہیا نکرتا س ےک ہیں و تہ تہائیں۔ 

مرکیان کے ساتھشادی میاہکیممانم تک علت وکمت یہ ےکہ ریگ ملرائو کاو مردہوںپاعورت +ائ ا ال اوران 
ا محرکی رف :اس ط بن زندکی کی رف بلاتے اوراس بودو ہاش شکی طر فآ مادوکرتے ہیں ج وشن مکی طرف لے جاتے وانے 
ہیں ۔ اود یعلت ج رق خی رسلموں مکافروںہشڑکوںء بی پائی ای ہیں اطر ان مر ین مم بھی در رام الال ے- 
وہ پٹ ہوک ہضردریات دیفیہ یش ےی ضرورت دن یکا نیا رکر تے ہیں ان کےا ال دخقاکدہعونہکافروں ہہ رکوں کے اعوال 
عتاتریں۔- : 
کفوڑکاح کےحرنی فوائرواسہاب 
نو اضالیکی,چمفی می باسلیسں دیائش پائی انی ہیںہ دو درا ایک ابت اق لک شا ہیں جاک اں او راک پاپ 
ےشرو ہوئ یس ۔ال کے باوجوطوغ انسای کات موں چیلوں اورکنیوں می ںایم ہوجا ناایک فطرکی ام رتھا۔ اہر ےہ پودے 
رو زین پر سار انساقو ںکا ایک مخاندا ن2 نہیں ہوک نوانسل موم کےساتھ بےشار خماندانوںل اورک خمائدانوں سے 
قریلوں اورکنو ںکاوجود یی ؟ لا زکی ام رتھا۔ ای ط رح زین کےمنلف خطوں می ںآ بادہونے کے ہدرک خددخال مزبان؛اور 
رز نیش کے ابا ے لا موال ہاش ایک دوس ے سےتاف ہو ناب ی تھا اور ایک لے کے رٹ والو ںکوپا هر یب اوردوردراز 
کےخلوں کےر بے والو ںکوان سے دورترر ہناخ ی تھا جا کہ چوایک دو ۔ ے کےکر جیب لیا دہ ایک دو ۔ ے کےر ف ار اورمعاون 
و ددگارہوں اود ایک خائدان ایک بردارگ ایک تیاور ایک ق م کالوگ لکرمضترک معاشردقائ یل تا یک دوسرے کے 
اتی ایک دوسرے ک ےی خنواہ اور ہعدردین' کر ہیں شاو بیا وش بھی ا تقیق تکومعت بات گیا ادریلوں او رکنہوں میس بای 
روادار کی بقاکی خاطرمرددورت شی یا کے دقت ا کا فارکھا اش ریو کی زبان میں ا یلوکن مکی ہیں ۔ پیا کو ہرپہلد 
یکم لک ےکی ش یت ن غکن کاب یلا طاکیاے۔ 
. کغارت م بجی ددع کارفرماہےک ایز ند کی خیادا نے امور ری اۓ جس سے انان اورک مر ہآاداورشادکام 
رہے۔النئیل اور بے جوڑشادیاں گا ای دب با یکا شی خی غاب تےکرلی ہے۔ برای شادیاں ہودلں کے ال ز و راو 
شر ے امیس جا اھ کرد یق ہیں اود بیگود تک یت گا موت ے- ۱ 


ہم لے تا ہی ںکیگورت مر دک درمیان اع اگ ایک شھدای ورس ی خواہشا تک یگیل ات وس وہای 


گرا تی دو عق ہےاضچائی الفت درف تع ہے دو رق رآ نگ مکواو ےکر زیاشوئی یم رش ےک ائیتفوای 
ام اس بت اورالت وراشت پی اتا ہےادرعد ٹاہ جیورت کے دل ی جھجاتش ہرک ہو ےکی ہول- 

















فیوضات رضویه (لشثم) 

(ابن ابد م) چہاں اب ام رکا امکان ‏ ےک کا فروں موھج فچ سس 
نگ ادر اد وا ئل پراٹ لیس گےء و ہیں ا ام رکائھی کان ہ ےک ران تعلقات سے ان کے خاندان اوس بھی متا ث ہواور 
طااب امکان ا ام رکا ہ ےک الیےنخلقات زنا شوکی سے ان واتما لک ایک ایی چون مرکب ال یگ اراس خماندان مل 
روش ا گی ےی رسک خواوکتادی بین رک ریگ راسلا می ط رم نکر نےکوتا ش۔ 

جو وص صاحب ان ہو وپ اپ جذہاک کو نکیوی رخ مو لہس نے تکاس گرا 
ال کے انان ش سکفروارقاداور بے د تی وب خی ردان چڑ ھھ او رر الا ایک رم ین نا یں چنا ہوجاۓے 
ش بجی ا کےایما نکا تقاضامجی ہونا چا ےکہدہاپنے خاندان انال اوراپنے دبع وا خلا تی ءاورعتا رواپ پرا نی 
جذ با تکتربا نکررے ۔ایے بے جوڑہ جوڑے ماد دا مال اوردین وا خلا کی ماہی اور خاندان اس لک پر با یکا مو ج بھی 
وت میں اودہ بال اخرت اوررسوائی دروسیا ی۲کاباععشپگی ے- 








۰:8 


فیرضات رضریه (لػم) (4۲۷۹ تشریحات حدايه 





ذکاات پنیا نع لک نی مطابقتکابیان 
علامہاہن ہام معفی علیہ الرحم ہت ہیں ۔ مکائ مس دکالت بیج ای کر ولا ی تک ام ہے ۔اسی سجب کے بی نظ رمصنف 
نے ولا یت کے ا کام کے وکالت کے بیائن ٹل ا نھ لکو ہا نکیا ہے کوک وٹ کی طرح مک لک تر فبھی نافذ ہوتا اذا 
اک اعقبار سے وکیل و لی ہوکاسے لہذا ا کوذکریھی خاندی حیثیت کے ساتھ ہے کیک ابوا لیم میں ا ال بجی بنا 
سے۔اس کے بدا کے سوا نز فضولی سے تلق اجیام انکر کے۔(مّالقری ئ ےل ۸ھ٠وررت)‏ 


اک ون کے ما شراورویل ہونےک ح 


ہےر ود7 کدورسے 


وَيَجُوْزلابْنِ اعم ان 


۱ ا٭ژُووسوسی ا 


عق یز تّيه رکال رك لامور ون آینٹ 





روج بِنْتَ 






مَرٰاهلِلزَّجْلِ ان يُرَوْجَھا يِنْ تفم فَعَقَد بعضرَة مین جا قال کر وَالشاؤمی 


الْمَراةُ لِلرجُّلي آنْ ۲ 1 
ْ لا يَجْوز کور .لهمَا ا را جة لا يَوَرْاَىيَكْرْي گا مَمِلکا ومعملہ گا تا فی الیع لا ا : : 
تفم می لی ضَرْررَةَ؛للَهلا ره یڑۂ ء ولَصَرُوْرَةً فی حق ال کل 
ولا ا الیل فی الیگاج سیر معز الام فی الْحفُوْقِ دزن التغِیْر ولَتَرّْجِمٌ 
الْْقُوْق الہ تلاف الیم مار عتی رٹ افو یوما تی ره 
َقَزلۂ زجج یَتَسَمَن الشطْرَیي فلا يَحتَا یج لی القبْولِ ۔ 
تمہ : 
اور (عودرت کے )کے بے کے لئ می بات جاتز ہےکردہاپے کی ا شادی اپنے سات ھکر لے ۔ام وسف 
فرماتے ہیں :مہ بات چائنیل ہے۔ج بکوئیعحور تی مردکو ہیا جات دےکرد ہا لک شادی اپنے سات ھک رتا ہے او رب 7.7 
ھرذد وا ہو کی موجودگی می کر ن ےق مہ بات چا ہوگی ۔ امام زفراورامام شالق خر ماتے ہیں: یہ چائزیس بوگی۔الن دوفوں 
را تکی دلیل یہ ہے :ایک جیٹس کے پارے میس ینوی سکیا جاسکتاک وومملک (ککیبت شی وین دالا اوریتکک (منن 
یت می لوالا ہویکتا ہے جیا کیٹ یدوفروشت مل بھی بج یم ہے۔ 
تام ا ش ای دی کے بارے میں ریف ماتے ہیں :ا کا سو جو گی ضرددی ہے کیونک اس کےےعلا و وکوئی اور فا نمی سکرسکتا 





یت نے 








فیوضات رضویه (طٹ) دہ 
ابدوگل کےعن مم اہ کی ض در ت نیس ہہوگی۔ مارک دی ىر ہچ ام یی رکرنے الا ہوتا ہے ادری متا اور 
ناقات تقرقی ہش ہے میرم ہاور دی توق اس (وکیل کی طرف لوم ہیں ید ےکامھ ال کے مخلاف ہے 
یدگ راس ملورت بی دوخود یکا ممگرد ہا ہوتاہے یہا ںت کک توق اس یکیطرف لو ہیں ۔ جب دوددطر فکادائی ہکا ا کا 
یق ل ذوشت( یم نے شاد کی دفو طر ف کین ہوگااوراں کے لے قو لکیضرورت یش ہوگی۔ 
کات کا کے جوازینتی بیان ' 
علامہ اب قرامہ دح ائش کیچ ہیں۔ "عقد لاح می ایباب بقبول کے ل ےکی دوسرے ووکیل بنا چاتڑ ہے !کیو یکر 
صلی لعل یلم نےع رون امم اوراہدائ خکواپنے اح می قد لکاوکنل بنایاھا اودلل ےچ کم کی اض ردرت ہے یڑ ہو 
مسکتاہے وی ددرحکیروکرشاد یکر اتا ہو چہاں ا کاچ الکن رد یکووکیل ہناسکاہے . کیک کیل الع ےم 
نے ام حی شی الل تھا عنہا سے میا کیا ام جح شک سرز ین بیس . طلاق یع اور جو ادرظا مآ اکر نے کسی 
دوس رےکووکیل نان چا ہے ؛کیونگ اس ضردرت پڑحکتی ہے جی اکرش یدوفروخت ش می دوسرےکوونل نایا جا تا ہے اسی رح 
انا مو ری کی مایا جاسکتاہے۔(كنق(.( 52ا ) 
شا گی دکالت ‏ سوا وش نڈئیس _اغیرکواہوں کے وک لکیا اس نے _ا اد یا ہوگیا۔گوائوکی ول ضردرت ہک اگ 
انگارکردیاکرٹیش نے چموکووک لیس رتایھا تاب وقالت تاب تکرنے کے لیہکواہو کی حاجت ہے وت نس یکوویل مایا 
کت جضین سے چا میرا جا نکر در ےق کیل خوداپن ٹاش ا ےیل لاسکنا۔ نی مرد نے عور تکوویل نیت وکورت انا 
نیائ اس ہی سکریی۔ 
مکل وم کہ کے نکاح وکا تکامیان 


ظا الہ فی گلھت ہیں کہ ج بی مرد نے عور تکووکی کیا کت اپنے ساتدمی را ا کرد ناکورت نے مرکو ۱ 


کی لکیاک میا فا اپ ات کر نےہأ ن ےکہائیش نے فلاں مردل مو لکا نام نےکر) یافلائی حور تل( موک کاام نےکر ) 
سےاپناحا حا ہوگیاقو لک یچگی حاجنتأڈل لس یکو وی لک یاکرفلالٰ عورت سے ات مہرپمی رانا کردے ۔وکیلی نے ام ہر 
پراپنا ناج ال گورت س کر لیت سی وکی لکا مکاجع ہواء پر ول نے اسے می ےکور رک دشول کے بحدرأ سے طلاق دے دک اور 
عو تگذرنے پرموئل ےنا حکردیاق2 موک لکا فا چائزہوگیا۔ < 

ٹل ےکہائسی عورت سے مبرا نیا کہ دمے ای نے باندی س کیا نر ہوا۔ لوٹ اتی بالف ما تال دی یا تا یلین یا 
بھی ہ ےکردباء جن کا ریو ہا فا بج ندہوااوراگہ پان ای ےکیا تج ہے۔ وی اکورت کے کٹل نے ا یکا حا 
اپے اپ یاییے سےکردیا جع نہواد۔ عورت نے اہ ےکا موں میس تص رفا تکاس یکو کی لکیا۔ ال نے اس وکا تک رنب انا 


۲ کی ا رھ ہی 






: [( فیوضات رضویه (لاٹ) 
ئا ےکرلیاہگود تکڑتی پے می نے خر دوفردشت کے لے کل نایا ءا کاو لف سلکیاتھا تو ماخ کان +داکاگھ 
نیا کاوئیل ہوتابھ تا ےکب انقیا رھ اکرا نے سات نا حکرنے_ 


ول س ےکہافلال ورت سے میرا فیا عکردےء ال نے دومرئی س ےکر دا یا و س ےکر ےکوکہ ٹھا بل ےکیا 5 


٠‏ باندکا ےکر ےکوکہاتھاآ زاذکدرت س ےکیاء تنا مہ بتاد یتال سے (یادہبانحاءاعورت نے فکام اون لکردیا ا ال نے 
خی رکفو ےئا کردیا ان سب صودرقوں مل ان ہوا۔ عورت کے وکیل نے ا کا لیا عمکٹوس ےکیاہگردداندحااپا اسچہ 
امت و از ہوگیا۔لونی رد کے رکیل نے انی انی پا جنوغ یا نبالغدے ہیا حکردیاپ ہوگیااوداگرخوبصورتکورت نے کا 
کر غکوکہاتھاەاس ن ےکا یمٹشن س ےکردیا یا )انس مق نہہوااوراخڑی ے یا حکر نے کے نی ےکہاتھا کیل ن ےآ کیددالی۔ 
کردیات تچ ہے ۔(مالیری اب وئ) 
قاحدہذکالت الن چیزروں میس چامۂ ہے چہاں اصل موک کے ای را سککاس کا متعرد برا ہی کے 

وکالت ان چیزدں یس چان سے چہاں اصسل موئل کے خی را کا مکامقعمد پور ہکا ہے۔(الف ردق )ا کی وضاحتے 
ہے ۔ کک عبادات یا متاللات می ایی بھی اہکام ہیں جہاں اص لآ دئی کے موا گرا کا وٗل اخ روا لد کی طرف سے عطا 
کردوطاقت کے مطاِن استعا لکرے مق ش لیعت کے مطاق ا کی ا ہے۔ ا اوت یی ہے۔ 
' ولا یضار کاتب ولا شھید (الخ) 
تس یکاتب او رگواءکوفقتصالن نہ پیا جاۓ ۔ا لآ یت شی یدبا نکیاگیاہ ےکآ پش س کتاہ تکرار ہے ہیں ا کو 
یداو باتک او اویل بنار ہے ہی ں لہا ا سےتکلیف ٹپل جاۓ۔ : 
جس طر نک کودواہا کی طرف سے ول نایا جا تا ہے اوردودواہای کہ پراترارثا عکرتا تا ہما لکاافتیارصرف 
اقرارنک ہوا ہے کہ پور ے دولہاکے اکا م ےپرد گے جاتے ہیں- 
تاعدب ردخلضصک متص اص لیس ٹین موکل کے فی رو دانہہو سے 
ہل جص سک مقصد لن شی مکل کے ہرازہ ہو ءا می وکالت پان ۔لاالفردق )ا کی وضاحت ے 
ہ ےکن طرۓ نماز می شک ینف کوک لی مایا جاسک تا کیو ا ظر نز اصل متصمدبیفذت ہوجا ا ےکرنما زکا مقصد بندگی اور 
کا فوع خضوخ کانکہارکیا ہے بین ول کےضنو ضوح سے موکل مس ددیقیت پیش بکق- 
یعرش مکھانےکاموابلہ ےکوی مکھانےااصمل مطشاءومتقصد یہ ےکس مکھانے ولا ات دو ےکی صداقت کا 
اہارکر اشن دوس رٹ کین کھانے سے پیل کی صداقت کا خجو تی لک ۰ 


سی طرح اشدضرورت کے ای زشبار کیل بھ کسی دوس ر نٹ سکو وی نویس بنایا جاسکتا رض نما الا ت و 











فیوضات رضویه (یلٹم) ٢(‏ 4 
واقعات اورضرورت کے موقع لن ا ا سکیل بھی وکیل بانے کے اک ہیں اوداسی و یھی ہی ہ ےک ہگوا وک صداق تکااتبار 
یں ہدکن کن او سحصی کیپھی انیس بجی ےکی ش ریت کنا ہوں سے دی ہے ساور یمان مج رکیل دنانے 
کامطلب ہیر ےکیشرکی طورپرایل اب تکیاجائۓے جوا کے جیادی متصمد کےخلاف ہے۔(الفروق) 
اخچار: : 
چقودگی زار حدودوقراص کے بہت زی و کل ہیں جا ں یکر یں مایا تا سادرنی عدددکاا ذو لک یر 
سے ال پر جار کیاجاسکتاے۔ : 
ایا جازت کے اخیرفلام اکٹ کےےشار یکرن ےکا 
َال ر رَتَِيخْ الْعِْد و ون مَوْلامعا موقر فان اجار المَوْلی جَارٌء وَاِنْ 
رَكَهتَطل ء رَكَدَك کو رَوََ رَمْل اْرَاةَبقر رِضَاھا آؤ رَجَْايقَْرِ رِضَۂ) رَھذ 
عِسْدنَا فی کل عق صَترَین افُسُولی رَلَه مَرْقْرفَ عَلٰی الِجَارَة .رَقَالَ 
التافيی سُا الَفُشُويی کُليَ تَطلَةهَۃٌ الد رو ِکیہ . وَالمُسُزنْل 
َفوڑ عالی ات اکم لو .وکا ا رک تصرف صَتَرَینْ یم تُشَائ لی مع 
زا صَرَر فی وہ تبَْية رر تک رای الین بَّة رد می 
رم ۱ 
0 ایا فلام او رکنیٹرکی شادکی لان دوٰول کے؟ تا کی اجات کے بی رموقو ف ار ہوگی اگ ر1 قا الکو جا ما قرارد ینا زی 
درست ہوگی اوداگرمست کر دیتا ےت ال ہو جا گی ۔امی رع اگ رکو یش کسی عورت کے سادا کی رضامنری کے ایر 
اد کلاپ سی مر دی شادی ا کی رض مندکی کے کردا جاے(قا ںکابھی میم ہگ )۔ یہار نزدکک ہ ال 
کی وجہیہ ہے :ہردوخق شی خی ریش ےٹتخلق موق متیلنش لکواس باتک ایر ہوگوواسے چ اق اررےوووقرنعظزر 
ہوجا ےگا“ نجنا جات پم رقف ہدگا۔امام شاف فرماتۓ ہیں :غیرتھاف٠ٹ‏ کے تا ترفات با ہوں گے اس عق 
ای تک وج سے مقر رکیاگیا ہاو رخیمتھاویأٹس ا سحکر کاب یہی ںکرسکتا برا کال مٹو جا ےگا مم کے ہیں 
تصرف کارکن اس کے الٹی سے صصاددہواہے اوروہ ای لکیطرف مضاف ہے اوداس کے انعقاوی روگ یں ہے ایی 
لیے ریمنعقد ہو چا ےگا لیکن موقوف ہوگ یہت کک ہمگرمتولٹ اس می ںمصصلحت دیج گان اسے ناف کر ر ےم او رش 









پنقید یھ 





فیرضات رضویه (ملٹم) 


وق ت اعم قد سے موخرہوتاہے۔ 





2 
77 خرت جابر بک بدللہ سے روایت ہ ےکن یک ری صلی الف علیہ و لہ یلم نے فر مایا جوخلام اپ مان ککی اعجازت کے لخیر 
یا حکرےدہزالی ہے بیعدیٹ ضس نک ہے۔(جائ تی نا الد ٹ۷۷۴۸) 

خلاماود ای یک کا مو کا اجازت پرعوقوفد بتاےءدد چا رکر ےت جاتز و روکر ےت باشل ستواوبع یں یا 
مکاحب یا ام ولدیادہغلام شس می کا پوت آ زادہو چک اود ان یکو جو رن ےگا ا کا ما لک موی ےگ مکاح اورشس 
پا ندب یآ زادہوا ےا نکوجوم رت ےگاپھی کا ہوگا۔( فا وکی خاش ءکتاب الیکا ) 
تصرف کے اقرار میں فۃ زانی بن یکا لاف 

امام شاف میف رات ہیں: رز ش۷ ڑم کا تصرف اط قراردیا جا ۓےگا۔امام شاننی نے میریل شی کی ہے: ا 
ایک عقد ہے اورخقراس ےق رکیا جا ٣‏ یکنا تکیاجا کے جج فرمتازخش سح مکو غاب کر ن ےکی صلاحی تال 
ہونی.۔ال لے اس کے کی ہو تے عق پا نتر فکون فذ کر ےکافا ند ہوکوک یی ہدگاادردہ با لت راردیا جا ۓگا۔ 

ااف نے ال کے جواب میس یہ بات بیالنکی ہے :تر فکارک اہ شش سےصادرہواہے تصرف کا ےق دہ 
عاقل ہے بالغ ہےاسلمان ہے اورا سکنبدت اس کے لک طر فک کی ہیی دحا ان کک یاگ اہ جوا نر نےکا 
ایل ہے اورصلاضیت رکا قذاس کے انتقاد کےالد روگ لیس پایا جانا بجی وجہ ہے :چم نے یکم دیا ہے یضعقہو جا ےگ" 
لن موتق فعور نت ہوگا ہا ال ت کک جب معلقہ یس یں میں صسلوت درک ےگا نان افذقرارد ےگا درضراسے مست روک ررے 
۴ ام شافق نے یلیل ین کی :عقوت راس لن ےکیاکیاہےاکرددسرے پیگمکو غاب تکیاجا کےاورخی سانش س کول 
ا سم مکو غاب تکر نے کی صلاضی تنس رکھتا ےا لئ ا لکاکیاہواعق با لکردیا جات ےگا تاس کے جواب میں مصنف نے 
بات میا نگ ہے یہ بات درعت سے عقرکواس لے لوک گیا ہے کرس ک ےع رکا یت کیا جا س نپ اوقات الیا تا 
ےک مق پیل ہوچاتا ہےاورا اکم دیس لاگوہوتا ے۔ جارخا ش ما کے اندیش روما طور یرود منعقد ہوا جا ےن ا کا 
ماس وق ت تک نا بیس ہوتاج بک خیار بای ہوتاسے اورسقلذ سی ای سور تکواختیانہی کر لتاد 
اییاب :قد لکیا ںتلف ہو ےکاگم 

وَمَنْ َال اشْیَڈو! آی قد تَرَوَجْت فَلانَة قَلكَهَ فَاجاؤٹ قَھرَبَاطِل ء رَإِن قَالَ احَرْ 
اشْفَڈوا آتی قذ رَرَمْنه ین قبلھ الْعَبزفَاجاؤث جَازء رَكَذلكَ ِنْ گا الْمَراً 
می ایی اٹ عَییع كلكَ) رَضدًاعِة ای عَیلقَةرَنعَمو :ریرحت :اق 





لے __١__‏ ام صه ےہ :۔؛ر م, 












رد ا 


کر 


ِن لان آؤفُطُوَِاِِن حجایب وَاَِيا بن حَانبِ عِنْنهُمَا جِلاًا لہ . 


0 


کا نے فلا کورت کےا شاو کر ہاو گرا گور کو کی اطلاح لے اوروہ 
اسے چا ئڑقر ارد ےق ہل شا راک رکوگ ننس یہ یی :تل ککوا ہو جاک نے اور ت کی شادک فاٹس کے سات کر دی 
ہے اد برا گور تکوا لکی اطلاح لے اوردہ اسے جائمقر ارد ےتوہ چائز ہو ۔ ای ط رع اگرعورت نے می بات گی ہوں (ت 
بھی می یکم ہوگا امام ابوپیاورا ما مہ کے نزدیک ہے۔ااممابو لیف فرباتے ہیں :جب کوک عورت انی شاد کسی خیرم جود 
شس کے اموک نے اود مر وکوا کی الا لے اور وو اے چا نتر ارد ۓ ویج تہوگا۔اس پٹ کا عائصل ىہ ہے :ای ىی 
خی وطرف سے ول یئوس من سک بای کطرف فو اوردوسری طرف سے اصیل نی من سکا۔یبان دوفو ں تففریات کے 
دیک ہے یکا مامماو لیس فک راۓ ان لف ے۔ 

شر 

وی نے لیا کیا اور م گیا ال کے مرنے کے بع دن کی اعازت پر موق ف تھا ار لانے اجاذت دک ہوگیاگر چ 
دوڈوں رف سے دض ولیوں نے ایاب وقو کیا ہواو زنوف نے کی ہوق اس کے مرنے کے بعد جا کنتی کرس نضو اپ 
سے ہو ا کو کرنا چا انی کرسکناہ قول ے ٹن کرسکنا لا کے می نے نے کردبا, ٹل ےل أ ون س۷ 
شا لئودت کان کردا پان ہاو کرو لان روگ را از ت جا کردا کے بعدموٹی نے 
کو لیارگی ور ت ے ا اکرد ےہ نے الد تک مو ےڈا نکیا پا ا دارم 

نے کان 7ں 
فضولی نے پا رگورتوں ےا ایک عقدی لک یکا اح کردیا می نے لن سے ای ککوطلاق د یدک ت ہاتتوں کنا 

کی اجار ت ہو اور پان عودقوں سے تفر ق قد کے رات ئیاح یا ارہ کان ش ے پارکاتیا کر نے او رای کک 
تچھوڑدرے۔(عالگیری) 
کور ٹ مر ادرف ریی؛انرنیٹہ یکیفون وخیرہ کے ذد بی نیا کے اکا عدالتقی ما 

عراللتی کے ذد لہ ثفائ کی مرہجضورت ہے ہ ےکہمردوزن رشٹرار کے ال کا نامہ بی دح طگردیے میں :قافو اح 
مضعمقدہونے کے لیے بای یجاب و '* دا نکی موجو وگ ضردرکی خی یئن کی جاتی ہے 

ش رم اس طرع کاخ منعف نی بح وب ذرلیقین قو تگویائی رھت ہق ضروری ےک زبان کے ڈو لیذ ای ب وقیول ہو 


. ہے نے بات سو 











فیوضات رضویه (جلاا) 

وو رسلران مر ایگ مرداوددذگورٹس ہیی تگواان موجودہوں ؛اگررجسٹرار کے پا ان دوفوں شرطو ںکی کیل و چائی ے٠‏ 
ب07 3 ہوااوران دونوں کےاز دوا گی تعلقات علالِ ہوں گے ؛ ور تہتعلقا تہترام ہوں گے او رکاج فاسد؛ گر دنو اس 
بھی نے ایے فاسدعلیقہ ہنا حکرلیا تاس ےکردو با وگواا نکی موجووگی جس ایاب دقو لک کے نا حکودرس تک ری یں 
بھی رجٹرار کے ذرمی ہلا کا مر یق اسلام کےتسور فا عکی وم کےخلاف ہے اسلام چاہتا ےک ہنکاح اعلاحیہ جو ءا گی 
زیادو سے : ود شی ہواودلوگک زوین کے درمیان علالی و چا زط یقہ نی ازدداٹی رشن ےآ گاہہوں اہر ہےکعدالق فیا 
کی مر جیورت ی اگ رذ الا یجاب دقبول ہو جائے اورگوا ا نکھی موجودہوںء جب بھی سی مقصد اجکی نی ہوکی :ا 
یصورت یا کے تھام یی اعکام غابت ہوں گے لن اگ ربکا فاسد ہوادرمردنے اس عورت سےصحب تک رجی کپ 
عورتکاخاندالی مہ ل2م پش ) اسےاداکرنا ہوگا؛ یزاس سے بہ یداہ جاے ذاش پیکانس بھی اس مردسے خابت بوگااوردد 
اس کے یر قرا ا ےگا :الیل کےکواس مردے میراٹیس ل ےگی۔ (جدیٹشحی کل ) 
تخرری ما ۷ن کک م 

تر کے ذرییگی نا ہکا گر یرددیی ہےکرطرفین یش ے ای کک جانب ے یا کیتلیتکاز بای اطبارہھ 
اورصرف ایک یطرف یتر میہو؛ فو لیت کا اظہاردوگواہوں کےسات کیا جائے اود ون گی ا گواہو ںکوسنادگیا جائۓ ٠‏ 
خلا زیدہ ہند کو ےکی ن ےت سے ات مب پنیا کیا ہندوکے پا جب پترییچیٹذ ال دودوگوا ہو ںکوطل بک کے الکو 
تح ربرسزادرے اور پچ ر کی ےک میس اسےقیول کرقی ہوں :اب ثکاح عق ہو جا گا؛ اکر ہندہ و ورپ ےک گواہو ںکونہرسنائے لہ 
صرف ای قولی تکا اظہاران کے سان کرے پازبانی اظہارکی ججاۓ صرفت کید دے اوداسی پرگواہوں کے ذتت اکر انے 
پاگواہیں سے بی زکراے ان تا ہسوتوں یش ٹا نیس ہو گا (د یی ال ) 
یفن سےذرییریوں گانقیض مم 

صرف لین پا یجاب بقو لکل ہؤگاء اس ےک ایک تو دو ںکیچٹس پا لک لخقلف ےدوس ر ےگوابان :فرش نکی 
ات پ رک ٹیس کت :ات یصورتلگن ےون کے ذدبوکئ ایک فرل وا کے لی ول ناد ےاودد کل 
و وا ہجو کی مو جودگی میں ہتیشیت وکیل ایا ب وقبو لکاف رض اضجامدے :لا نرہ ءز یکو گی فو نکرد ےک میک مکوائس با تک 
بلیل بنائی ہو ںکری اپ نے آپ سے میرا ا کرددہاب زی یکر ۓےگردوگواہو کی مو جو دی یش کی ےک یتم لوک گواہ وک یش نے 
فلانہ شٹ فلال ےکا 2 ەکر .7 شاب ہو جا گا اھ دی ےک گوہان ا لئورت سے واتف اور تارف ہوں رشن 
اک دم ے وشیا کاوکیل بڑانے کے ہا ایک فی سیوا اویل بنادےاوردوسرےف ری کے سائے یت ویش 
اکر ےاوردوس فرب قو لکر لت بی بح ضعقدہوجاے ۔(جدیشخی سال :فا دق ال ) ۱ 





ا ےر ےر ۔۔ہ٭ تت۹[ ۔ تا 






فیوضات رضویه (جاٹم) لص 








مر گی۔ عمش وک ے نے ےکو۔ ہے وو ےد سو رد ےگ ک ہے سے 
والطلاقِ والاعتاقی عَلی مَال .وَلَهُمَا ان الْمَوْجُوہ شَطر الَقدِ ؛ لا شطر خَا 





مر عص ےم 


فی الع لاف الْعَمُوْرِین الْعَانیِن ؛ لان یَنتقِل کلام لی الْعَاقدیْن ء وَمَا 








جری بَيْنَ الْفَصُولَِْ عَفْ تام رَكَذا الْخْلع وَاتَهُ :نَا تَصَرّك يَمِيٍ يْنْ جَایی 
کا رھرے کر سے 
تی يَلژُم یم یہ 


ہرم 
اوداگ رمق چاری ہڈورفخویوں کے درمیان ا پھر ایک فضذلی اور ایک ال ٹف کے درمیان' وبا کے مطاان ‏ جائ 
بھگا۔امامابو یف پیفر اتے ہیں :روٹس دو طرف سے ماود وین فذ ہو جا ےگااو افو ہق موقر ف بواہر 
کی مال عطق ولیک ادا شی کے ادخ مآذاءکرنےکا رم ہہی۔ان وفوں حراتکی یل ہے :ھچ 
مو جود ہے دو ق ایک حصہ ہلا حاض رہونے کے اطتارے مقکا ایک حصہہو جا ےگا ورای طرر ری جوف سو جودے دہ 
تی عق کا ایک حصہ ہے او رکا حصآ یگل سک ک موق ف یں رتا لیے ال ہوگا۔ 

جیاکہما لک فر وخت شی ایماقی ہوا ہے لیکن دونوں ططرف ے ما مور سپ ا مال کے پرخلاف ہوگا روا یکا کلام 
خقدکرنے دانے دووں فریقو ںکی طف پیل ہوا ےھ چزوونخویوں کے دریمیان سارک ہود مل عحقد ہے اىی طط رح ضع کا 
تعلم ہے با ا لچیی دم رصورٹ ںکٗ ام ہے چوکہ ال صورت میں مرداپےزق اھر کرد ایا یہا ںت کک یہلا زم ہوجاۓ 
درا کے ذد یکل بھی ہو چا ےگا 
دکالت نا یس شرائا جز دی کانتی بیان 

جب یہ باتا چیہ بتاد گن ہےکہ ٹا کے وی لکوہیا انی ںکردددوسرے ہے لگا ہڑجوالدرے۔ ای اگرقورت نے 
کی کید اکا جھ کر ےاتقودر باب وکیل دوس رےکووی لکرسکا لن دوس رے ے برحھاسک ما او راگرپظو ںکو 
عردیا ارت نے ول با ان مل ایک نے ٹا حعکردیا چا نزنہیں۔ 











فیوضات رضویه (جلٹم) 
جو سویڈ ہے کو وی لکوا سام وا دا 
وو گرا نے وکالت سے مز لکیاق ج بتک وکی لکوا سپاعم نہ ول نہ وگا ا یڈ 





نز ہواتھا ءال نے نا حکرد یا ہوگیااودکرمردن ےکی خام کورت سے اح اوک لکیاتھ پچ رموگل تے ا کور تکی ماں اہی 
یا حک رکا دکال تح مُا 

بس کے کاٹ چا دنر مو جود ہیں ال نے مکاح کاو لکیا تمہ وکالت مل ر ےکی جب ان یس ےکوئی اشن جھ 
چائے لس وق وک اپ دکالت ےکام لےکناہے کس کی زبان ہو ای ےی نے و چا تیکیلڑکی کنیع اتل 
ہو چا فو ؛ الین کھاہال ہا + ال کے سوا جو زہکبااور کیل نے وکا حکردیا کچ نہ ہوا۔ (عا گی ری ) 

لام شر این شا کی نی علیال رع کھج وں_ 

اگکرکوئی نس دوول جانب سےفشوی ہو الیک جانب سے نول اوردوم تی جانب سے اسیل ہو اوک ادگ ہوقان اردں 
صورتوں میں مکاح موقوف نہ ہوگا گیا مپن عم اورایا مھ کے نز یک پاش ہوگاء مم لوف اس کے خلاف ہیں ان کے ند یک سے 
مرقوف ہوگاجت سر ای ک فو کی طرف سے اییا بکودوس افو قو لکر لے ال اق موقوف ہہت ہے :قولہ(ا سکاقل ) 
کہاگ چردوکلاموں سے ایاب وق لکرےہ میخلاف ہے ال کے ج برای کےٹہض حواشی اورکای کی شرع ٹس ہ ےک انھروو 
کلاموں سے اس نے اداکیا تذ الا تھاقی ناج مووف ہوگا ءالکو یس روکردیا گیا ےکیونک نت انل کے خلاف ہے اوراس قی رکا 
اعحاب رہب می کوک جو یں ے۔ 

اگرلٹڑکی بالقہ ہوق اس سے اجازت ناضمر وریی ے یی ین ون و 
ری یا نیا کے بحدائل نے رضا مندئی ظا ہرک تذ امام پصعم اوداماممتھہ کےقول رفا اح تہ اونگ مہ بال کی مو جودی می خوہ 
ا کی رف سےنضوٹی ہےلہذ اددفوں اماموں کے نز دیک رفا موقوف ن ہوگابلکہباٹل ہوگا اہو :او راما ماب لوسف کال 
پر چان ہے۔اضاٹی عبارت عاشیشائ یک ے۔(رقارءم ٣۳۲۷ء‏ یرت ) 

علامان جا من ی علی ارح ہک ہیں۔ 

اگ اڈ نے یکک اک می را یا کردے اورک شی نکی اس صورت می اگرام یٹس نے اا کا تح خوداپے ات 
کرل ان چائزنہہوگا ۔( نت القرر وج <بش۱ے٣اءطوریضویگر)‏ 
ولیک کاہدایت کےخلاف :کا حکردانےکابیان 

طَمَنْ سَر رَجْلا ان بُرََجَ اْرَلََفَرَ ج جۂ افْتيْي فی مُفدولم رن وَحۃۂ 


و عو وی کو 


ها4 للا َجْة !لی تيذْهمَ لِلمعَالقَ لی الد لیذ فی اِخْذَاهْتَا غَْرَ 








عَمٍْ ِلْمَهَالَة ولالی التغیینِ لقم لی ین الَقرِیْق ۔ 


طےصلےلے__ ‏ مم 











فیوضات رضویه (جامم) 





ا 2 
اوداگرکو یش کی وکیل سے يہ سی کسی ورت کے ساتھ رانا عکردادوااووکل ایک شی عق مل ا کی شاد رد 
عدقں کے ساتمکر واد ے سی ایک بھی ا کا لیا نیس ہوگا۔ان دوندل کے :اذ ضہہدن ےکی وج یی ہے :و وو کرد 
اتا کےخلاف ہے اوران دوو ‏ ودقول جس ےی ایک کے۔ بھی اس یس ہوگا ونگج طود پر یہ با یتین کی 
جاقاورنجی پت اسان یش سے پلک کے ات ہواہیہناتف یلاہ جا ےگا۔ 
2 
جب میٹ کیا کرفالی ے می ریہ یکر کیل نے کرای ےا مکردیاہوگیاادراگروکیل ‏ ےکہا فلا کی 
سے میرکگ کردے ای نےلڑاکے باپ سالک جھدے لی ت کہاگ اب وک لا می نے اس نڈ ے 
اپنے میک لک نا مرادیا تھا 2 اکر کی لکا لف نی کےطو ھا اورلڑکی کے با پ کا جوا بھی عقد کے طور پر تھا تو زائر 
بوااو راگ جواب عمق کےطود تھا ق میا :یگ رکیل سے ہواموکل سےتہبوااور اگ وکیل اورلڑکی کے باپ یل مکل ےثار 
ک تلق بات چمیت ہوک کے بعدلڑکی کے باپ ن کہا نے ایلرک یکا کا اع پوکردیا بی کہا ری سے ول ےیا 
می سے ہیل ن ےکہائش نے قو لک ولک کیا اس وکیل سے ہوگیا۔(عالگیری ) 
وی لکاکنن رکےسات نیا ںکرانےکابیان 
فإوَمَیْ امَرَه ایر بن برَرَجَه امْرَاةً َزَرَجَة اَنةَِْرہ جَازعِنْة ابی عَيْقَة4 رُجْرعَالی 
لاق ادلَفط َعتم ال وکا الج زز ال ان برَرَجة تقو ر1 انلم 
یَتَصَرَقْإِلَی لمْتعَارَفِ وَهُر التررُ با ُا فلت المزث مُنَْرَة اَؤمُوغغزٹ 
عَمَيیٌلَهبَسْلَع تَا .رَذْکرفی الْرَکَ لاو ضر الف وین ھذا الیضتاۂ 
تشم :َو ايل زی ازم بلق 0زج لگاٹ الائیمنڈنی 
زی بالكءِ ء وَاللَه تلم . 
تَْ ۱ 
اک روش سی وک کو انقیاردےکہ دی عورت کے ۔اتھا کا شاد کرد ےو رکیل ا کا نا اک یکن کے رھ 
کرد ےقامامابوعیفہ کے دک یا جا ہوگا۔ امام ابوعضینہ کے :یک اف ام ] و“ مطلقی ہےاورکوئی عم تب نہیں ے۔ 
امام ابو یف اودامام گجھفرماتے ہیں :یہ ایس ہوگا ینہ راس صورت می جا ہوگا جب دہ ال کا نیا ںکفو می ںکرے۔ بے 





ےہ بجہ 





فیوضات رضویه (بلم) 

بے ہیں :ا عرف می تا جو رن مشترک ںیا 7ا چا ینار یی یاضلی مک ریا جا پھیعرف 
میں اس ئورتکاآ راد جونا زی لآ ۔اا تن کاب الصلل یس وکاقت کے باب من مہ بات ذکرکی ہے :ئل صورت ۱ 
می کڈ وکالیا :کنا سان کے یف ہے جوان دوفو ں رات کےز ر رک ۓے کیکیکوئی ین اس بات سے عا نہیں ےک 
و ہمطلق شاو یکر کے وی کا تھا ای لیے حا لکیاگیاے ہک ا حکونوی کیا بے ۔ اتی ان تال مترجاتاے۔ 
عرف دعاد تک یتم رذ ف: 

وہل جوبار با رن ےکی وج سے لوکوں یل پہوجاے اورد وکا میم الفطرت شی ای لوکوں کے ہاں مقبدل وپیندید دہ 
(الغراضش۳۷) 
ع فک اقام: 
عر فک تماقا ہیں۔ الٹرضعام اسر ف نام ۴مف 
١ا‏ ۔عحرف عا کا ات یك : 

والفا ظط جن کےسعالی خرف(عام معاشرے ) جس متوارف ہو ں اگ ران الفاظا کے وولغوئی معالٰی کے مطابق ہول یا 

نہہوں اہی الفاظط کے د+معانی مرادہوتے ہیں جوعامملوکوں یں بچانے بات ہیں ۔ 

ان کی شال بے یتین کیا دوجس رین لکھاۓےگانق عرف عام یل ان سرک سے مرادک رکا یا گا ےکسرک ہوک یا 
ووسرئی جوا ساشرے می دا ہواو شس بازاروں مخ یدوفر وخ تکی جائی ہےاگ راس ےکبوت اڈ کی سرک ککھا یت ایام 
نیس ٹون ےگ یکیونک ام ماش رے می لکہوت ا چڑ کی سرن کی خ یددفردشت با کاکھا نا انگل رای ہیی ۔(اصول شاشی ) 
۲ حرف فا ص انت یفن : 

وہ الفاظ جوکسی خائص شع بافن ءطبقہ ماگردہکی اصطلاح ہوں وہ الطا طاعرف خائص کے طور بر اتال ہو تے ہیں جیسے 
رٹ سب اور تج لا ۓے نوا تکی اصطلام ٹس اع راب کےطور پر استعال ہو تے ہیں جیک ان کےاغویی مع یکوکچو ہک رتو یو ںکی 
ماس اصطلاع بن پچگی ہے اوراس اصطلا سناب نات فو رااستاذ کےکلا مکامطظا وق رب ات ہیں 
۳ عرف شی کانش یمن 

دو اصطلا حات جوشری اکم کے ساتھ خائ ہوں اس وجہ سے ان کےلوی مع ی کون کفکردیا گیا و اور یل شرئی 
اصطظا حات کےطور براستعا لکیاچات ہو ای مال جیلو وصوم ءزکو2 ور وغیرہ کےلخوی محاٹ یکوپھوڈ کر نکااستعما ل ری 
اصطلا حات یش عبادات کے اھ خاش ہو کا ہے اب جب بھی ان الفا کو جانا یذ ال سے ماد خائس مات ہی +ولی 
یں ضکبان ک فو سعانی کی طر فقو کی جا ہے۔(ل خاہ) 











وی ہک ہے 





فیوضات رضویه (جلٹم) 
عرف ٹیر نعل قکومتقی دک رن ےکاوالنئیں ے ۱ 

اگکرکرئی عا مکی کو ہد ےکر ے :کسی قورت کے سا تم ری شاو کروو! ایرد کیل ی دسر ےئ کیکیر 
کے سائتق اس ح اکم کی شادٹیکردئے امام اوعضینہ کے نز دک اپ اکر درست ہوگا' کیو افناعور تہ ملق ہے۔ائی طرئ ول 
ن ےکیگ کیا دوسر ےک کے س تھا مکی شاد قکی ہے ناس پر جم عائذْی لک جاس کرک نے اپ ال ذائرے 
کے لے الیاکیاہوگا۔ سان : کے نزو یک ایی اکرن جا نزیس ہے۔ائ لکی وجریر ے :مشلق لفط سے مرادد وضو مہوت کے جوکرف 
کے مطا ہوادر ٹرکد وصورت شی مرف کے مطا ای موم ہہ ہوگاوو کٹل ای حا مکی شاد سی الیک ان کے ات کرے جوا 
حا مکیکفوہواورو نوک زازثورت ہق ے۔ 

ا الما نوع کی طرف سے رجواب دی کیا ہے :عرف کے اتقبارے اف ظا مہو مشترک ]کی عا روا بجی ےلوگ 
آ زادگورت کے ساتٹھی شاد یکر لی یں اورکٹروں کے ات بھی شار یکر لیت ہیں ن2 مضتکصورت می ای ایک پیلک 
ایا رکیاجاۓے و درست ہگا- ۰ 

زوسری صورت بی تی ہے :ال سے ماد فی ہواورایی عرف مل نکومتیٹڑ سکرسکنا۔ یہاں مصنف نے ہہ بات بین 
کیا ہے :ا ھن ےکتاب' امو کے تاب الوکال یس یہابت ذکرکی ہے :صامجن: کےنزدک رگم ہمان“ سے بل 
ظر ہے کیوکیشادی کو یپ کرک ہے۔ شادی یش وی لک ردام لکرنےکامقصتصرف بی دو شاد گنوم ہو 











لام باب برکے جیان یس ہے بچ 
اب کبیا مطابقتکایان 
ولس اب نہووالہا ری ض فی علی ارح کھت ہیں رمصنف جب کا ارکان ادرشرائا اح سے فا رر ہو ئے میں ذ اب انہول. 
نے می ۓٹتحلق اجک شع ہکا شرو ںکیاے۔ہ کے دجو بکانمایط رح ہے نن ظ رر عقدکادجوب ہوتا اہ ایرد جوب اور 
٠‏ ادا گی می عق رکی شل ہدگیا۔اودمبراس ما لکوکتے ہی ںکو کک مع کے بد لے میں دیا جات سے اورا کی شف الفاظ استمال 
ہوۓ ہیں۔ان می پننش در جع ذ یگ ہیں۔ 
وََُ امام :الھُر ء وَالصَةاق ء وَالْخْلَةُء وَا٢َجْرء‏ وَالْقَرِيصَةُء وَالفر, 
(خایترحٗابداي ٣۶۲٤ء‏ وردت) 
نم تر فکامان 
یع بدالشکن بج مو یگ ہیں ۔اصطلائ فق یں مبراس ما لکوکچے ہیں جوعقد ماع کے بحدکورت تفع حاص لکرنے 
کے پر نے دیا جا نہے۔ یکین مقہاء ٹےکہا ہے ہہردہ سے جو کک اع کے بد لے یں تو یکو دیا اتا ہے ۔ البہاس کے مال 
ہونے می ں نا فحقیت ہے۔ . 
فا رٹواٹع نےکھا ےکہمہردہ مال ہے جوا سے بامباشزت سے یاخاوند سےتقق زوحیت سے جبرکی ود پردم سے 
پانے پاضلع کے بکھوٹی(مگوای )سے واجب ہو جانا ہے ۔ خر ہب ارہ م۵ ۲۶ا ءاوقاف باب ) 
قرآن کے مطاب نع ممبرکامیان 
( انَمَا اسْتَنمَششْم یم می نوم أمورَهْنَقَربصَة وا جُنَاع عَليكُمَْمَا 
تَرضَیْمُم ہن تد الْقَرصَة ا اللة گان عَليمّا عَكيْمًا ۔(النساء )٣۳۰‏ 
جن کورتوں سے نیا حعکرنا چا ہو ان کے مبرمقررشد انی دواورقر ارداد کے بع رھ ر ےآ یل میں جورضا مندکی ہو 
جائے ءاسی می ں کرای ۔ بیکک انل (عز ئل ) علم وکمت دلا ے۔ 
(۲زافوا النْساء اه رٌّيِعلةً نطب لكُم عْ مَیْمتلمتفت فَكُلزهُمَيتَا 
مِیت ۔(النساء )٥۰‏ 








فیرضات رضویه (طجلشٌ) (۳۳۲ 
او گر ںان کے مبرختی سے دو پچ اگ رد ونڑنی لی ےا یی سے ید ےد ےکا ك اکا 
(٣(‏ لا جْمَاع عَلِیْکُم ان كَلَه الا ء ما لم تَمَشُوْهُیْ و نَفر ضز لهَنَ قرِنصَةً 
َتتْمْرْمْیٌ عَئی المزیع فتزہ نی ایر َتزہ تَا بالفزْفِ عَكَّعَلی 
الْمَحْيِیِیْنَ ۔(البقرہہ٢۲۳)‏ 
ت مال یی اق ور ںکوطلق ددہ ج بک تر نے نو اھ نایا ہوا مر مت رکا ادا نے بر ےکورور 
مار پہال کے لاک اورک دست پراس کے لکی پ دستور رگ کی چو اجب ہے + بھلاتی والوں پ۔ 


ہے کے ومک 


ر۳ ین کَنفْمزْهی بن قبل ا تَمسُوْمیٌ وڈ لَرَسْْم رش قیضف مَا رضم 
لان م_مْمْم از یَنقرَ لی يد غفتۂ اہنگاج رَآَغ تعُْوَا قرب ری ولا تْمَرا 
الْفصْل َْتَكُمْ اك الله یما تَعْمَلُونَ بَیِیْرٌ ۔(البقرہ+ے ۲۳) 
اذ گرم نے عودتقو ںکو اد نکانے سے پیلرطلاقی دید اوران کے لیے ہہ مق کر یے تھا تنا مق رکیا ا سکانرف 
داب گر یےکیگورتی ما فگردین یادہ زیاددادے جس کے اترم وکا ںکیگکرہ ہے۔ اور اے مردو اآھارازیاد+دیا 
پ یزار سحذیاد وفزدیک ہےادرآ و شی ۸ا نکر نا نوا بے ئک اللہ (عزو٘ل ) تھا رےکام دکید ا ے۔ 
احادبیث کے مطاإ یگ مب رکایان 
() یسل شریف می ےہول کیچ ہیں نے ا اون صد یق یی اللہ تھائی ما ےسوا کیا خسل اد 
تائی علی یل مکام کات فرمایا : حضور( صلی ار لم یم) کامبراز داع مطہرات کے لے ساڑ صے بارواوقیتھا اشن 
وہہ دینے۔( تچ سلم "کاب اشائ اب العداق) 
:۰ )۲( اپوداودوئسائی ام امن اح رشی ار تال عنہا سے دراوئیکنجاشی نے ا نکا یا نیصلی ار تھائی علے رم 
۱ کے سا ھکیاادد ار ہنرارم رک ےتضور( صلی انٹر قالمیغم) کاطرف ےخودادا سے اورشڑعیل بن ض تہ شی اللہ تعالی عن 
کے ہم راو ھی ستضور(ضلی ارڈر تال علیہ لم) کی خدمت می ئگ دیا۔ زس نکی ,رق۶٣۳)‏ 
(۳)ابوداددور مدکی ضائی دداری راو گپرائڈر بن سعودرضی ایر تائی عد ےسوال ہوا اک ابص نے کا حکیا اور 
مہ ریں ہندبھااوردخول سے پیل ال لککااتقالِ ہوگیا۔ این مسعودیشی انقر تعائی عننےفرمایا :حور تکوسینشل ےگا نم ند 
زیادہ اورالس پرعدت ہے اور سے میراٹ نٹ ےکی ۔معفل بن سنان ای شی اڈ توائی عنہ ےکہاکہ مرو نت وانقی کے 
پارے می ول اللہ ملیااللہ تھی علی نے اییاحیگرفر بای ھا. یی کراب سعو دش اولہ تعالی عغل ہوۓ_ 
(باح تزك۷۷۸۰) ١‏ 














فیرضات رضویه (ِمم) ج۸ی 


(۷) عا اک تی عقببن عام شی اللہ تائیٰ حر راوی 1 تضور( صلی اولہ تعائی عل لم ) نے ف میا :یتور 
ہے سان ہل( مض رکف مرل الد مت )۴٤۹۷:‏ . 
پرنددتے پر شیدکا ان 

دا برای نی سن کے سات ھی رتسب رش لق تا عن سے روایت ےکور( صلی الہ تال عیب م) 
نے فر مایا :جیٹس نیا کر ےاورفیت ہے ہوک گور تکہب رش سے پھوندد ےگا :ننس روز مر ےگا زی مر ےگا اور سی ے 
کوئی ےت بے اور بیفیت ہوک ہقجت ٹل ےس یرد ےگا فو نس دن مرےگا ئن رگا او رخائن نا ری ہے مہ 

( نشرک ۷ابس ۳۵ ءرلم الد یٹ ۰۲ے ) 
مرکو کر بے لخی رفا کے جوازکابیان 


رَیَمِے الیْگامُ 


ا 





اؤہ را4 :رو الیگاع عفد یا وَازدرَا جِلَة 
تح باررْعَیْي ‏ تم الْمَهرُوَاجبْ درا قرف الْمَعَلِ یهت جال ِکرہ 
ِگمة الیگاج ء رکذ اتوه بشَرط انل مھرَيَا ِا بَا : ینہ لاٹ می 





مم 
تورٹاب درست ہوتا ےکر چراں یس مر تی نکیا گیا ہا لک وج یہ سے :لخت کے اعتبار سے لف مکاح کا مطلب 
انام( ئیۓے )یا ازدوارع (شادٹی ہونے )کے قد کا :ام ہے اود وو زوین (میاں بیویا) ےگمل ہو جاجا ہے ۔ بش یت کے 
انار سے مب رواب سے برا لگ لک عمزت دا تا مکوظارکرنے کے لے ہے اس لی کا کے درستہ ہونے می ائ سکاکر 
رن ےکی ضروتٹنیشس ہہوگی ۔اسی طرع اگ رکو گیٹ عورت کے سادا شرطیرشاد یکرت ہےک راس( عورت کومیرنیس ےگا 
(فو دح درست ہوگا) ا کی و رہم میا نکر پچ ہیں اس میں حضرت امام ما تک علیرال حم کااختلاف ے۔ 
کی اد گی تا پت تر جماتکامیان 

حافظائمادالد ین کھت ہیں۔ 

جن کورقوں ےق اد داٹھا ان کے اس فائدوکے مقا بل یش مردےد ری ےاورآ یت میس ہے و کیف تاخذونه 
وقد افضی بعضکم الی بعض لی قم مرکو رقوں ‏ ےکیےلد کے عالا نہ ایک دوس ے سیل ے ہواورف رمیا و اتوا النساء 
حصدقاتھن نحاته عورقوں کے مپریوشی دےداکرواورتف ایا ولا یحل لکم ان تاخذوا مما اتیتمو هن شیا لا تر 
ج پوگودقو ںکورے دیا ہوا می ے واپش ینا تم رام ہےەا ںآ یت سے کا مت پرامتقدالا لکیااہے پیک تد ایا ماس“ 
میں ش روم فھائیکن پچرینسوخ ہوگیاء : 


سے 




















فیوضات رضویه (بلم) 4۲۸۳ ۹ 
انام ش ای اورعلاس ےکر ا مکی ایک جماعت نے فر مایا کہ دومر ص ماب ہوا پچ فوخ ہوا ٹن سے ہیں انی ےبھی 
ڈیادوپار ا اورضورخُہواء 

اون کاقول ہ ےک رف ایک بارمباح ہوا بی رفس وخ ہوگیا 007 
ضرورت کے وقت ال لک اباحت مد ے+ 

عفر تماما یل ےی یگ ردامت ای کم رد ام نبال اب : نلحبسعیر: بن ھب راو رہ دی اے من 
کے بعد لی ال سم یک ق رات رد ہے اہ فرماتے میں با یت نات ہک باہت نازل ہو ے٠‏ 

ین جمپورال کے خلاف ہیں اورا کا بہت بن فیصلہ ار ذس مکی حضر تی والی ردایتکرد یق ہے جس می ےکر 
ول ا شی لعل مک نے خبردانے دن نا سے اورک یگیٹوں کےگوشت سے ف ادا ال حدبیٹ کالفا کپ 
اکم یں مقر ہیں یسل شریف ٹس ححفرت سی رہ بن معدجنی ری اف تقال عنہ سے مدکی ہ ےک مک کے نز دو می ود 
آفنرےیمل مڈیم کے سا تھے تھے ب نے ارشادفر ا ےلوگوٹل نے ہیں گوروں ےط کرنےکی رخصت دی یار 
چیک ب اشجارک متا نے اس قیامتکک کے لے را مکر باہے جک کے پا ا مک کوک عورت بوق اس چاہۓ 
کا جچلوڈڑ دے اورقم نے جو رجھکیس دےرکھا ہوا بل سے الع سے پھ لو مل شرف فک ایک اودردایت بل ےک 
آ پانے تناد دا بل بیف رما یاتھاء بعد بی کی الفاظط سے مروکے۔ 

. رٹم یاکتقرر کے بر اگ رق بدضامند کٹ ےکرو کوئ مر نی ١ا‏ گے جک حعہ مو لکرنے والے زا لکایے 
مطلب جیا نکمہ لت ہی ںکہ جب مدتمتقردوگزرجاے مد تکو بڈھھا لت اور جود یا ہوا کے علادہ او رپچھ دہ می لکوئی گنا 
نیس دی سک ہیں1 اکر اہ پیل کےمقررہرکے بعد جودے چکاہے وقت کش ہونے سے بشتر رکہد ‏ ےکم ہیی ات اتی 
مدت کے لے لر ہکرت ہوں پچ 1گ راس نے دی مکا پک گی سے پل دن بڑ ال ےت جب مت دی ہو جائے ق را سکاکوئی 
دبا یں دوگورت نک جا ےگ اور بک ھک راپتے رت کی مفال کک لے الن دوفوس یس مرا ٹ نیل شہبیکورت ا عردگی 
وارٹ نہ ہپمرد ال گور تکاءاورجمن رات نے ا جم وشیا مسنون کے مہ کی کے مصدا نکہا ہے ان کے نز دی فو مطلب 
صاف ہہ ےکا مب رکی اداٴگ یج یمان ہورہی ہے جیےفربایاہہر۔ با سمافی اود بجی دے دیا اکردہاگ رم کےمقرررہوچانے کے 
ادشورت اپے دا یکو یٹھوڑے ےت نکچوڈدےصافکرد ےی سے دست پردارہوچا اذ میاں بیو یل ےکی پہ 
کوٹ یگناڑیں_ 

ححضرتہتعخری فرماتے ہی ںک لوگ اق اردینے ہیں پرنکن ‏ ےکی ہو چا ۓ وا ور تاچاتق تچھوڑد ےا چان :امام 
ابن ج رای ای قو لک پیندرکرتے ہیں_ 
رت ائن با فرماتے ہیں ماد ہ ےکس ہک ول دی پیا کے جوا ےکردےپھ راس نے اورا نک ہونےکاپہ را 















[ فیوضات رضویة (جرر) (ہ 4 
پوراافختیاردےء مر ارشادھوتا ہ ےکر الیم یم ہے ا ن کا کا می ججوعلت وقرمت کے تلق یں جورنتیں ہیں اور عحنیں 
میس ایس دی ہف لی جاتاے۔(نفی راب نکی القر:٣۳۴٢)‏ 
یر ھےکردوق ہہ ری نی نراہب اریہ ۱ 

حعرتفاق حضرت بن ستودکے بارے مم نق لکرے ہی ںک ان ے یش ک تلق پچ اگیا یجس نے ای کگودرت 
سے نیا حکیا درا لکا مت زی لکیااد برا نے ابھی دخو نی سکیا ایی ذو اچی ہیدکی کےساتھ ماع کیاتھا اور دخلوت 
ری کہا لکااتقالی ہوگیا جحفرت ان سعودنے ای کگہن تک اس منلہ ہرور جنگ رکیااو ہچ راپیے اج بادکی فیاد پرفرایا 
کہا گور تکودہ مب رٹ گا جواس کے یندا نع کی عودتقو کا ہے لیشنی اشینخش گی ید وکا ردیا جائیگا) نداس مم کو یگ سوگانہ 
زیادتی اودالگورت پیش پرکی دفا تک عد بھی واجب ہوگی اور لکومیراٹ بھی گی ۔ ری نکرحضرتممتقل بن سنان انی 
کھڑے ہوے اور کینے گے کن یکر صلی الشدعلیہولم نے ہمارے خاندا نکی ایک کورت برورغ بیت اش کے بارے میس می 
محمد یا تھاجوااس وت آ پنے جیا نکیا ےنعقرت ان سحودری بات دنر بہت نشی ہو ئے۔ 

(ت ڈری ابودا وف ائی داری )معگووشریف: جلدسوم:حد یٹم 409) 

حضرت این سس موکوائلہ تزالی ےلم پشل ذپات وذکاوت اورد جم وف راس تک دولت بی فراوالی کے سا تہ عطا تر بای 
تھی بھی ایی ہے ےکوی بے نا وقوت اہتجادکے ذد اع رح فرماد نے تےک دو کان وحد یٹ کے پالکل مطاِق 
ہوتا نہیں نے اپن یقت اجتچاد سے ا لا شرتی فیصلہسنا پت2 ایک صھالی حضرت تل نے علی الا علان بی شبادت دٹ یک تخرت امن 
مسعورک یہ فیلہ خحض ری لی ایل علی الم کےعم کے مین مطابقی سےکیوک ہآ تحضر ت لی الل علیہ وسلم نےبھی ام یحم کے ایک 
محابلہ مین ایا بی فیصلہ صا درف ما تھا چنا خی حقرت ان مسعودنے اپٹی ال جات یہ ہت زیادہخوٹ یکا اخھارفر ما این تی نے 
می ر ہبی ف مائی اددمی ابی فصآ تحضر تل ال علیہؤعلم ےم کے مطائ ہوا۔ 

دہ پالا من یی تعرستدیی ادرسھا کی ایک بتراع تکارۂ لک ت کال عصورت می لعورت عدم دخو لک وجدے ہر لق 
داز ہہوثی اں اس پرعدت واجب :ول ہے اوراے شو ری میرا بھی لق ہےاس پارے می ححضرت امام ش اتی کے دوقول ہیں 
ایک عفر تی کے موا ے اور دصرا ول ححفرت ابی حور کے مطا بی سے تحضر امام انم ابوطیق ہاور ضرت امام ات رکا 
ملک دی ہے جوحضرت این سعودنے جیا نک ہے- 

میٹ نے سکیتے ہیں۹ م تل کورت کے ا ہبرک کے ہیں جواس کے باپ کے ادا نکی ال گود تو کا ہو جوان جا وس بل 
ال کش ہو خرہ ال ءز مان تفلء دیندارکی: ارت دش بتکم واوب اوراخلاقی وعادات۔ 


۱ 
٘ 













فیوضات رضویه (بلكم) 
مہرکےعد مت کیرک صورت می نگ یکایان : 
علا ان ق ا شی رم ال کیج ہیں ۔ہہرسعلوم ہونے کےعلاو جا نیش امام شاپ یکا صکک بی سے پل شر 
ہے :شی ا کاعل مو چا ےکرکتناہے "پچ رک ہیں :اورایط رم پرا کا جس کی مقدار ول بو با کا حول پچھول بی 
ری اختاف کےا کا ہوا یں ۔(امی نے بش ے۹ اء وت ) 
ماکاک مد رکایان ' 
رفا ا معدارایاتا 





لن عق شرع خر هار يتَ رف الَعَلِلمنڈر نال عَمر رم الَنرا 

اسْيذلَاّا پیصَاب السَرٍق ۔ 
تم 

مرکم از مقداردیں ددہم ہے۔لام شاف مات ہیں :ہدوچ جوسودے یقت ب یکن سے گور تکا ہر 
بھی م کت ے کیک گور ت کا ہےذاا ںای نچ یعورت کے پردہوگا۔ ہار دی بی اکر لی علی کا 
مان ہے:أدں ددم ےُ میس ہوگا'سا لک ایک وج ہے :ربوتکا ہجو واج بکیایا ایال 
تل کےعزت وا را مکودا جح کیا جا گے۔ اذا ا کا انداز ہا نز کے مطاب ہوگا جوصاحب حییت ہواوردوکم اک یل 
( درجم ) ہے اودر ا کا الال( یا قباس چورکی کے نصاب پرکیا جا ےگا۔ 
تی اتیل 

موق زدنیت عااہل ہونے کے اس مواوف کو کچ ہیں جوگور تکواسی کے شوہ رکی طرف سے دیا جانا ہے ۔ ہکےہ 
دی غیت نمون ا ک ےت ہد ےک ایک شیا ہے شی رو۰ ما کے وتت بیغ کر ےکہہد بای نہ جا گال 
کا نا جا نہوگا۔ ا کے وقت م کاذکرکر اچ ہونے کے لے ش ٹس ہےاگ رم کا 1کر کیا انز ا کی ہو جاۓ 
گا اورش ہ یرم پزشل واجب ہوگا_ 
مکی مقدارییں نُاہب ار لد 
عائم نال سے روایت ہ ےک نےعبداف ین اس رین رہ سے ان کے دالدکےتوانے سے س اکر قیفر ,کل 
ای کرت نے دو جوتیاں مہم رک کے ا حع کیا تق رسول اوفیسلی الف یدلہ یلم نے ال سے وچ ایانم جوتوں کے بد نے میس 








[ فیرضات رضویه (ل) 

ای جان دا د نے داش وہ اکی نے کش کیا ال ٹ7 پ صلی القرعلی ”لہ یلم نے ا کو از تہ دے دتی۔اس باب ش 
حطر تپ :او رر گی بن سعدہابوسحید الس ء اہ چابراورابوعدرد ای سےبھی روایت سے عم بن ری کی حد یٹ یج 
یوےس سمش رر شس ا یں دی کر 


ہے۔ مفخیان کیہ شافثیء اجدہ اسواق کا بج قول ہے امام مالک رات ہی ںکہ مر ار دینار ےک نہیں اض (ن تا 


اطاف ای لکوڈفرماتے ہی کزہہرد دد ہم ےکی ہوا( جائع ت نی اء نال ۔خ۳١٥)‏ 

ش لوت نے مہ رکے ل لی ام مقدا رک نی نکر کے اے واج ب تر اردیا ہے اورنہائ کی زیادہ سے زیادوکوئی حدمترہ 
کی ے پاش ہرکی حییت واستطانعت پر وقوف دکھا ےکہ جن جس ق رم رد دی ےکی استطاعت رکتا ہوامی قھ رمترر 
کرےالبقد رلک ےک لیک حدضردرت ری ہے تاکیکو ٹل اس ےکم مبرنہباند سے 

نیہن کے مسلک یس مرک یک ےک مقداروں درہم (۷۷ء "0 امپادل) ےکرک یمر نے اتتامبرباندھاج 
یں د ری( ۹۶ ۶س گرام ند ) کی قجت ےک ہو مر انی ہوگا۔ 

خرت امام مالک کے دی کک س ےک مہ رکآ خرکی حدچوتھائی د نار ہے اورتضرت امام شانقی وععخرت امام اح بیفرماتے 
یں کہ ای رش نشی قبت دن ےکی صلاحیت تی ہوا کا ریا ندھنا جائڑہے۔ . 
ازواج مطظہرات اورص اج زاد لو لکا ہم : 

ام الو مین ححضرت ام حیہ کے علادوقمام از واج معظبرات او رتحفرت فاشمۃ کے عطاددتمام صا تزاد یو کا بر ہا عودرہم 
چا ند یکی دار۵ ے۵ اماش نشی ای کک ذ۳۰ ۵گ رام ہوی ہے۔آ پل کے نر غ کے مطااق ای کو ۳۰ کرام چا ند کی قجت تقر ما 
۸ور پے ہوئی ہے۔ام الکن ام یکا ہہ ار اور ہم ا ارسود ینا تھا چار مار در ہم پا رے برار چو ماش نشنی ار ےکلو 
ے گ۰رام چا ندئی کے بقدر ہوتے ہیں اور چا دی کے مو جودون کے مطا اتی ا لکی قبت ات ہزرارحخزن سواڑا لیس (۳۴۸ء ) 
بپیعأے۔ ‏ 

محفرت فا طز ہر ,کا ہہ چارسومشتا ل قرو تھا اس تال اتھار سو ماش شی یکلہ ۵ ےگ رام چا ری کے بفدر ہت ہیں 
اور چا دی کےےمو جودہنر مغ کے مطابقی ا لکی قمت ایک زار بای دو ییموثی ہے- 

ایند رچا مدکی کے سا قرو پےکی ب۔مطالقتآ ٦‏ کل کے دوریں درس تکال ےکیوکیہ پاکستائن یل رد ےک ت ہت بہت 
ذي باددکریچگی سے ال ہرذ مانے میں چاند یکا قر تم مکہ کرد پےک این کا نداز وکیا کناے۔ 


مر مقار اولہ راہب ار اہ 


عفر تل مین سح کت ہی ںکہایک دن ایک عورت رسو کر لی ووض علیہ مل مکی خدمت میس حاضر موئی اور یگ لکن ٦‏ 





فیوضات رضویه (مممخ) (4۸۸ 

ول ال( الف علیہ ںم) نے اپے 1 پکوآپ(م لی ۃلم) کے لے ہدیا کک گدتدی ککزٰ 
ری یہاگآ تفر تل لہ لم نے اک بات کاٹ جواب ضد ا دای آ پل لعل لم امش عی ےک بک 
حا یھڑے ہو تےاو رکش کیا کیا ول اڈیسلی علیہ لم رآ پ ا ئود تک خضرددتگسول شرکرتت ہول تال ے ہر 
ا عکر دیج ۔آ پ مل ال لیہ مک نے پ اک کا تبارے پا لکول ای یز ہے صقر ال مود تکو می د ےسکوانہوں 
نے عنت کیا اکسا تین کے علادہ یھ یس باند ھھ ہوئۓ ہویں میرے پا لکوئی او یں ۔آ پ کی لعل یل نے ف راب7 
کرک ڈمھڈ 2 اکر دو ےک ای می جب ال نے بہت خاش کیا ادا لوگ نی کی بر ےکی اط 
لم نے ان سے پوچھا یی ترآن شس سےکچھ اد ے؟انہوں نے عو کیا کہ ہل خلا خلاں سورس او یں۔آ بل 
العلی دم نے رایت رآان بی سے جو پ ہیں یا ہےاکی کے سب ملین تہارا نا للئورت س ےکردیا۔ اود ایک روایت 
میالفاظ بی ںک۔آ پ لی لعل دم نےفر ایا پا نےتہادا کال ئورت ےک دیا۔ لود ایک روایت مم بیالفاظ ہیں 

یآ پپمک علیہ لم نےف میا جاوٹ نےتھارا یا ا ئورت سےکردیاتم ا لکقرآ نام اکر 

۱ (فاری لم مفکد و شریف :جاسم :حد ینم 05ھ) 

7 تحضر ت “لی لعل نل مکی حوات ما کرٹ میک ارک خورت اپی؟ پک آ تحضر سلی ال علیہ لم کے لج 
یک ہا اد پ یلما کے رتو لکر لی ارد ہودت؟ خحفر مس اٹ علیہ نلم کے لے عال بد ہق 
یور پل یا علیہ یلم برا لکا بجودرداج ٹیل ہوت تھا بای کے لج نا پپمکی ال علیہ ریلم کے وقت می پائقا 
اورضاب چائز ہے ہیآ پ ال عایہ ٹل کے خدئ میس ےتا صرف؟ پک ال علی کم چی کے لے جانھا پان 
رآ نکر مک بآ متای پدالت لا ےو 

رین فورت ان( صلی علیہ م) کا ہیتگرد ےش سے کے ای حا سآ نا چاے ) اور 
کی ال لی و چھی اس ے کا اکر ا تدولدرت ال ہین ا ےگ ریا جازتعر فآ پ یکو ےساون 
کئی۔-_ 27 ٦‏ 

ا بارے مل انی نیل سی ہ ےکیترت امام شافقی کےز و یگ اخرہہ ر کے لفظا ہہ کے ڈد بج نکاح کا جوازعر فآ فضرت 
شی لم کے لن تا یی او کے لئ چا نہیں ے۔ : 

ج بکتفی سٹک یہ ےک افظا کے زربیرواں را سب کے لئے چا گرا صصورت ش الہ رکاواجب نہ وناعرف 
آتر لاف علیہ ذلم کے لن ا ہذااگ رک یعورت اپآ کٹ کے سے بیہکرے اوردٹش اسم کرقولکر ےت 
اکیاہب کذر می دوفول کے درمیان ثا ہو جا ۓےگااورا ننس پرموش واجب بدگااگرچردہثورت ہ کاکوئ کر یکر ے یا 
مراف دی کیو شرگر دہ ےلہذ اتفی مک کے مطابق مذکور پل یت کےافاظ رحَالِصَةثَكَ )39 سالاحزاب 50:) کے 


ہے موک مفید ‏ ےہ مر یں سے کے سے یو ے سے مر سے ےو کے ہار ںا 








٠ :.-.90‏ ے۴ جب ھی کس ےپ ےکی کر مو کر اس سے سے وہ 7 
[ فیوضات رضویه (یلٹم) ۳۷ک تشریحات عدايه ( 
مع ہی ںکراپےآ پگ یکرد ہے وال فور تکامبرواجب ہو ۓ ای رطال ہونا ضر فآ پل اش علیہ لم کے ہے 

(ودو خسادما من حدیدم (اگر راد ےکی گی ہو) سےمعلوم ہو اکا ڑم مال بھی امیا ندھتا جات یٹواودو 
تی یکم ترکیوں ن ہواشرطیہمرددشدرت دڈول اس پراشی ہوں- 2 
چناغیمفرت امام شی ادرترت امام اج کا بجی ملک ے اس بارے یس 1مم پش ابو ضیف اورتضرت امام ما کک ج - 
ملک ہے دوابڈداے باب مل ڈگرکیا جا کا تک دیل حضرت جا رکی بیردایت ےج لکودارشنی نان کیا ےکرحدمٹ 
(لا نک وا النساء الا الاکفاء) الو لکر لی ال علیہ کلم نےفر مایا عودتو ںکانیاح ان کےکغودی سےکیا جا ےگاادر 
عورق کا ماع ان کےو کر یں اود ددہم ےک مہ رکاانقپازکیش ہے۔ 
فی مک کک جا یر دالنی او بین ہی م مقول منرت ٹلی کے اس ارشاد ےبھی ہوتی ےک رترستجی نے فر ما کول 
ددم ےم کا می یں۔ 
حر ت کی لکی اس روای تکوضننیرنے ہیل و لکیا ےکی خض رت صلی ا علی بل ایم ول اک ہآ پ ال 
علیہ نیلم از وا مطبرات کےمقررود میں سے بپھ ھی الفو رین جا کرنے سے پل دے دتے ای ل جآ پل اللہ 
علی لم نے ان مال ینگ رفا ا کی کو بھی چ زخواوو ود ےک اڑیب یکیوں ض ول جا ےذ لےآ ‏ کسفکا کے 
برا گور تکولہ ر کے ور بر پوت رہ پور ےسکوں ابی ہنتخ علاءرنے بی متاخ کیا ہ ےک رثا کے بحداپٹی ہیوک سے اس وقت 
کک جا نکیا جاۓے ج ب کک اس کےہہ رش سے رنہ ہھاسے دے دیا جا - 
چنا ینفرت ان ع ال حرت اہ نپ رتفرت ز ہرک او رتخر تاد ہکا سی مس کک تا نکی بی ےکر جبعفرتگ 
نۓحفرت ما لے نا کیا2 آ تحضر ت صلی علیہ یلم نے یں نیت فا مہ کے پا ال وق کک جانے سے مانع تک 
دی‌جبک کک دوحفرت فا لرکوان کے م ٹیس سے پچھنردے میں حضر تی نے عون شک کہ ارسول الد اس وفت اذ میرے 
پا چھڑگیائیل ہے خضرتیسلیاوٹ علیہ یلم نےف مایا کرت فا کواپی رود دوتضرتہگی نے رت فا دای ذرودے 
ین تا پا اور یمعلوم نۓےکححفرت فا ہکا را رسومشقال پا ند یکا تاور تحضر تل اوذعلی دم 
نے ح تل یکواس مقررر دم رے ایک ذد ہکا یرد اعم دبا لہاان حخرات کے ند یک مقر وم میں ےکی الفو نیا 
جار تل پچودےد بنا واجب سے ج بکرحفخی کے پال بی تحب ہ وداج ب کیل ہے۔ 
حنیٹ کے خریالفاظ سے پظاہر, معلوم ہوا ےکآ یسل علیہ دیلم ن ےی رآ نکو رق راردیا چنا و نے 
اسے چائز رکھاے ج بکحخرت امام مم وین کے نز یک یا نویل ہے ووفر ات ہی ںک اس صورت می ٹشیا یتر7 نکو 
رقراردے کے نیا حکر یی کی صورت میس کات ہوجاتا گر خاوند رٹل واجب ہوتا ہے اور چہا ںیگ اس ردام تکا 
تعلق نار شاوکرائی (سما معكم ا ترف پابدل کے لۓےئشس ہے پکمسویت کے اظہار کے لے سے“ ین اس چد سے 








١ 





(قیعات عمق و 
معخا یی ںکق ران بی سے جو ہیں یا ہے اس ےسب ہن ےتہارا اب لگەدت ‏ ےمد اگ یگل رآ نکیاریں 
ای فحورت کےسراتھ ہواتھ نو تجولیت ا سلا مان کے نابح کاب تھا پرقر رکیل دیاگیاتھا_ : 
ما سکوق رآ نکی یم دیاکرو یمور جو بن تا بل یقاب تھا ہة ایا ال جا تکی دی ہیں ے ےکآ فضرے 
صلی لعل ںیل نے مقر ن کو رقراردیاتا۔ 
ریت کے گر یدن می نی نراہب ار بعر 
ححقرت اس بنا الک سےردایت ہ ےک دسول ایی الشعلی دآل دم نے صصفیہکوآ زادکیااورا نکی آذاد گی اناپ 
مت ریا باب مم تفر ت یہ تھی روایت ہے ہفرت ال کا دی ٹن ہے نل مھا کرام اویردوسر ےج تپ 
ا گل ہےامام شانحی ءاحدہ اور اسواقی :کا بی ول سےٹننس علاء کے تر ری کآ زاد یکم مقر کر انکروہ ہے انی کے ڑزر 
آ دی کے علادو مت رکا چا لان پہلاقول ذیادوش ہے۔(جائع تر ذری :نال ال یٹ:۷۷) 
پر مقداری أقری راہب ما نوا خواہ رکا موتف 
لم ازم رکے تیج سم یش ایک روای تل ہے ج ہم فی ہش ٹیش یکرتے ہیں ہل بن سعدماحدکی رش اتال 
ا ارت ہی ںکہایکعودت نی لی ان علیہ لم کے ال لاو کی اےاش تال کےرسولسلی ا مل رم ںآ پےآپ 
کو پ کے لے عبکرنی ہوںء نی ا شخلیہ لم نے اکا طرف دیکھا ادا ری اد وکرنے کے بعد ےک ری جب 
عودرت نے د یھ کسی ال علیہ ےلم ےکوی یھ را دو یی ھا ہکرام مس سے ایک سح یکھٹاہوااو رک لے 
ال تھالی کےرسولی٥لی‏ اٹ علیہ یلم اک رآ پا ئود ت یرود تل ۃ میرے ساتھا کی شاو قکردیں +رسول اکری مس اڈ 
علی لم نے فیا : تیرے پا کچھ ہے؟ ال مھالی نے جواب دیااےرسول ال کی خلا تھا ایا میرے پا بھی٠‏ 
یل العلی لم نےفرمایا ا وا گر دالوں کے پاس دکھو وکا ہے وٹ جاے ‏ دوسا کیا اودوائیں؟ سنا تم 
یس ما۔ یی ال علی کم نے ف ایا یھو گرا ہ ےکی ای یل جائے و گیا اددا آ یلگا ادا کے 
و لی اف علیہ مل ما کت لد ےک اگوی ھی کی اکن میرے پا مہ پادر ہے ای یش سے شمف ا دیتاہوں :وس 
ال علیہ یر بانے گے :ا یکا مک یکر ےگ رات ان اتال بر پھشی نیس ہوا ونس یل ا علی لم کے بات 
نکر یراد جب زیادودی ٹر پان کل دیارسول ا٤ک‏ ملا علیہ 1لم نے اسے جاتے ہوے دبکھا تا سے وائیں بلاتے 
ام دیا جب د ودای ںآ پ2 لی ال خی مرف بانے گلہ :کچ ےکنا تق رآان حفظ ہے؟ اک نے قواب دیا لال فلال سورو جن 
ہے نلیا علیہ کم نے فر مایا کے( ہنی ھ ھت دہ و نگ تی ا یسل الع بک مفرمانے گے :جاوی نے جھ 
تھی تر رآ نکر حفظا ہے اس کے بدلی یش ا کا الک مداخ لم ص من( ۲)5" 


۔. ےپ رم 











١‏ ذیرضات رضویه (ث) 
قایس حدیث می ہ ےکم کھی ہکا ہے اورزیادوی جس سے مالی حاص٥‏ لکیا چاسکتا ہو ملین اس میں خاوندادر یدک 
را منداشرددئی ہ ےکمدہہچہہیرداشیا ہو ای وا لکیہ شک الد کیاکی ہے- 
(ہام شاٹتی اورسلف ادبع۲ سآ نے وا لے جمپورعلا کرام رحم الڈ رتا یکا مجی ملک سے ۷ر یہ ہابوال ناد اب الا تب ؛ 
ھی بن سعیررلیث من سعدہاوراما تو ری ءاوزاگی سکم بن خالد این ای اورداودہ اورائل عد می نھا کرام رص الشِتعالٰ 
تن اورامام مالک کے اسحاب مم ابن وھ بکاھی می ملک ہے۔ . 
مچازیوں ء لع ربوں مکوفمول ۱ اورشامیوں وخ رہکابھی سی ملک ہ ےک رض پگ خاوداورہیوئی راشی بو ٗی چا دہ 
زہادودد ام رمشلاجۃا رد ےکی انی او ٹر ویر 
ہیں درم ےگ نکر ےکا 
روَنَرْسَفی ان عَنْرَْكَلَ لعَفَرڈ) اتا .رکال رکز :لب تھُڑ انل رت 
تل ےی تا لا بَصْلخ َھرا کایةایم رکا آّ کََاة ھذو الَسیيَةِيِعَق التُرْ رَقذ صَارَ 
لسَيً بَالَشَرَة ء گاگا ما حم لی ھا قد رَيَت بالْعَترَةِرضَاما با فُژنھَا ء 
. وا مُغتَرَ دم الّسےيَة ؛لنهَا قد ترْسَی بِالتمْليكِ مِن عَيْر عرَضِ تَگرمَاء ولا 


تَرْضّی فّہ بالٰعوَض الْمسِیر . 
ہے 


جے گر درجم ےک م رمق رکیاگیا ذذ ہوا رےئززیک اکور تکووں دبھ پیش گے۔ امام زفرفرماتے ہیں :ا ںاور تکو 
2 2 س7 الک وع ہے ج زگ رونے کی صلاحیت نہ تی ہواگراے ےک رلیاسائ تو زرکویادومعددم ہے۔ جھارکی دشل سے 
ہے: ب مل شمد مقدارشراجت کےتن کےاتقہارسے فاسد ہے ندال کے مد کےساتھ ہر درست ہو جا ۓگ ۔درکی دو بات جھ 
عورت کت نکی طرف لوق ے تقد خورت دو در ہم پرداشی ہو جا ےگ کیک دوس ےک یھی راشی ہیا بارے 
می لے شد زار نہ ہونے کا غبانی سکیا چا ارکب لوا تعورتعزت دا رام کے پیش فی وس کےف ری 
لیت نے (لتی وی نے )پراضی ەجال ہے۔اورد دا پاارے م ریھڈ ےکپ پرداشییس وی غَ 
عور تکا اکم م رر برداشی ہونے نی بیان 

خشرت با رک مک سو لکری لی الہ پل نے فر پا نے اپ ود کے مب میس سے چچحص لور تل 
دھیاظابں٣‏ پٹ رکرستو اججود ید یہی تا نے اس قور تکواپے لے عا لکرلیاہے۔- 

( اوراو وچ شر یف:جلموم: حدی ٹ ٥۸۰۸‏ ) 














فیوضات رضوی (بلامم) رقف تشریحات مدایه 

رت عام رہن زی کچ ہو ںکقلہافزا دک ایک رت نے ایک جڈی ول اکٹ ےا کیا تل رم 
صلی لی لم نے اکی سے مایا تم کی الداری کے ہاو جوا پکوایک وڈاجھل کے بد ٹ ےجا ےکر دی پرداتی ہر 
کس یی لس کے باوج یم خود لدارادر ایت خاتن ہدیا صرف ایک جڑاجوئی کے پدرنے١‏ پچ ےآ پک جوا نےکر سیر 
راشی ہو( ال ائودرت ‏ ےکہاکہراں یش راضی ہو ںآ پیل ال علی ےل نے یعا بل یما اتل -- 

: 727 تار کے ٹن نظراس ہدی ایی منٹٹل بیو لکیا جا ے اکن ا لک میتی زیادہ مناصب ہ ےکہ جب ال 

عودرت نے ایک جوڈاجومی کےکوض نا حکیا ا سکا اح ہوا درا اپ ہز کے مال کا حا ٥ل‏ ہوکیاجب دوال 
جوڈاجوتی پردراشی موی2 گیادداپنے ١ل‏ مس سے ایک جوڑاجوتی سے زیادہ ےت کے متبردار گن لہز او لکریم سو 
علی 2یکم نے ا ںکوچا رھ اود وہ ال صصورت مل اس کے چائز ہونے ریخا فی ہا لے ند ن ےم 
شافرد کے نکی کی دی گیسیوٹیں ے_ 
یں درم رہواورحبت سے کل طلا پادے دی جاۓ؟ 

رز َلَّعْقَ تل لْحْرْلِيَِ تب عَنْسَاَنْد فلت 0ل تی اللا, زیااۂ 

تب الْمََعَةٌ كُمَااذَا تم یس شیا ٍ 
تم 

گر ردلایا)عورت کے اتی تکرنے سے پپلرسےطلقی دیدے جار ےعلاء کا یک پا داد 
لام ہاگی۔امام زف رز یک ال مل سسا وس ماع د ینا اجب ہوگا جیا انال دق ہوتاپے جب ال (عورت )نے کول ہر 
مفررنکیاہوں 
صحبت ےل طلاتی دی ےکیاضصورت یں ہہ رکابیان 

ادا نشی ھت یں قد کے بعد ول ےچ طل ق کاو یا ماود اہ منضس رین نے فایاہ ےک یہاں 
مر * سس "سے کا ہے دخول سے پل طلاقی ےد ینابگہ کا بھی ابھ نیس ہو ورطلاقی دے وین بھی چا ہے ؟گوائل 
میاورت کے پاعدول کے ای لل عم ہےکہاپنے مقدو راس صورت شں مد وکورت کے ساتحوسلو کک را چایتے۔ 

تخرتائی نبا فرماتے یں ال کاائل حادم ہے اوراس ےکچ نکی ہے اراس کم پٹ اہے شی اگ الا از 
خلامویرددےاوراگفلس چا ھک ےک تج نکپڑےرے_ 

یی خر مات ہیں درمیاضہدرجہراس ڈائرہ چان ےکایہ ہےک۔کمحددہ شاف اورچادددے دے کشر فرماتے ہیں 
پا سوددہمدے؛اکن یر بنفرباتے ہی غلام دے یاخوراک دے پاپڑے لے دے+ 


تح 











حتطت 
[ فیوضات رضویه (بلثغ) ط( 4۲۹۳ تشریحات عدايه ( 

رت انان نے دل جرد تھےیان پچ ری دویوی صادہفر بات خی سک ا وب تو لکی دای ک مقا ہل 
تقر پھیگیائیں۔ 

رام ابویک قول ہےکہاکردہفوں ا فا ”کی مقدار یں از مکی تال کے نماندان کےمہر ےآ یی وق واوادق 
پان 
حرت ادا شا یکا فان ہ ےکک چیب فا نوز سکیا اسکن کم ےکم جس چی رک شف فان واوراسا بکیاجا 
کنا ہے د وکا فی ہوگا۔ یر ے نز یک ات یراہ ہے یق نمازپ انی جاک وو جائۓ ؛کوپہلاقول معفرت الام کا یت اک یھ 
ںکاکوی ند موی کن مہرےنزدیک ہزیر ےکرک ےکی ددجم ہونے چا ۔ 

ححضرتک ہایب نگ رسے مروکا ہے اس بارے می بہت سے اقوال ہی ںکہ پرطلاق ول یعور تکو نہد اسباب د ینا 
جا ہے باصرف ای سور تکوشنس سکیل لاپ تہ ہوا ہو 

چوس بکیلے سکت ہی ںکیوک ق رآ نکری ہش ہ ےکآ یت (ولسسمطلقت متاع بالمعروف) بب ا لآ یت ےم 
سےس بکیئے وو غا ہت کر تے ہیں ۔ اط رح ا نکی یل بجی جآ یت (فصعصالین امععکن) لین اے نلیا علیہ یلما 
وو ےوک کرت ارات دنا کی گی اودا کی ز یختکی ےا1 نہیں چجھاسباببھی دوں او یں اچھائی کے 
اتی چو روں میں یا از واج مطبرات یں ج نکام یی مقر رقااوجتضودسلی علیہ مکی غدمت م تھی ؟ جگرائیں۔ 

سعی بن تیر اوالعالی جن بصرییکاقول بجی ہے۔ ام شاٰ بھی ای قول بھی ہے اوھ گۃ یں۔ان٤ياارك‏ 
ول یے۔ ِ 

پا ضککتت ہیں اسا بکاد یا اس طلاق وا یکوضردری ےجس ے لوت نہ ہوک ہوگورنررہھ کا موی1 لن کرمحں 
ےآ یریسا ایهھا اللذین امنو اذا انکحتکم المومنات ٹم طلقعمو ھن من قبل ان تمسوھن فمالکم علیھن من 
غند.ةِتعتدونھا فمتعوھن و سرحوہن سراحا جمیام لچ اےایمان دلقم جب ایا دا ثورت سے کا ںکراویچھر 
یس تھے سے پیل اط تی دےدوق ان ہا رف ےکوی عد تی جوعدت دای تم ای کچھ مال اسباب 
دےوواورس٦ئگردار‏ ےچھوڑ دوء 

سیرین می بکاقزل ےک سور ا2ا بی یا یت سور یق وک یآ بت ےضو ہوٹی سے حفر تکہل مین سعداور 
اب واسیدفر, ماتے ہی ںکہرسولاڈی٥لی‏ ان علیہ لم نے حفرت ام بت شگیل ہے نیا ںحکیاجب دہ رقصت ہوک رآ میں اورآپ 
نے ابا ات بڑ ایال ذرگو ا نے برا ما ء1 پل لعل یلم نے الواسید ےر اپواسے دورگین کپٹے دےگررخص تکروں 

تی راقولی بے ےرعرفایصضورت میس لطور فان کے اسساب ومتاکاد باضروری ہے ج حور تکی ودام نہہو گی ہواور 
جج تی ارت ہوا ہواو راگ وخول ہ وکیا ہو ہم ملین نادان کے دستور کے مطا اٹ دیناپڑڈ ےگا اگرمقررت ہواہواو اگ رمقررہو پا 












فیوضات رضویه (۷ش))_۰ (٣۹پ‏ 
ہاو رخصت سے پیل طلاقی سے دے7] دا دا پڑےگاداکر یگ پچ ارد ینا ےگا وی اض 
ہگا۔ ال ال مصیبت ز دوقور تکیلے دہ ہے ننس سے ت لاپ ہوانہپر مقر ہو ادرطلا قہ لی _ 
جحفرت این گمراد جیا رکا یچ قول ہے وص علا ا یک وجب لا تے یل کہ پرطلا دای گور تک رون پچجورے و 7 
چا نے ان کے سوا جنر کے ہوے قرو اورتہ ماود بیو یکا نل ہواہوہمچی مطلب سورۃ از ا بکی الک یت رکاے جو 
ار سے پآ تہکٹ شی رٹل مان ہدوگی ہے اودالی لے یہاں اس خائ صور تکیے فرب گیا ےہا می اتی وصسحعت کے 
ماق د کی اور یب اپکی طات کے مطااقی رے۔ ۱ 
حفریشمی سےسوال ہوتاہ ےک یہاسباب شدد ین وا اک یاگر فآ رکیا جائےگا؟ 12پ ف ماتے ہیں اپ طاقت کے برار 
دےدےء ال یی 2 ال ہارےٹل اککوکرفائو لکیاگ یکر وجب ہوتلز 5ا لوگ ضرددا یک کت رر 
(ای نکش لبق ×سسں) 
نول ےک طلا قیصورت شماہہرکے بارے م۲ خی راہب 
ححثرت این سسجود سے ددایت ہےکران سے ا سک کے بارے مل یو چھا گیا ج شا عکر نے کے بعدم مق دکرنے اور 
عتکرنے سے ات بد چائے ین سودنے فرش ود ت کا ہر کے انا کا وو کے ما ر با۴ ارہ 
زادہ٤ددفودت‏ عدتگز ار ےکی اوراے ناونر کے مال سے وراش تھی سلہگیءاس بمنقل جناسنالن ءکھٹرے ہوئے اورقر ایا 
کرسول ال نے بر دہشت داش کےٗتعلتی ایی فیصاہفر یا جں' اک پانے فیملہکیا ےا بعر تئپرایٹریىسورین 
ہت وگ ہو اک باب شس رت برا ےنگ ردایت ہے( ئع تفر جلداول: حد ٹر ۵ة") 
مھودےے کی ےد یٹ سوڈم یا ادانی ےک سندوں ےم دی اض اد م60 
ایا پل ےمان ڈ رگا ات اورا اتی ءکا یی قول سے یس سا ہکرام اوردیرعلا کا ای کل ہے انہوں نےےفربیاجب 
کو ایا ارت سے ایا کے اوہہ رنفرر ہکیاجاۓ تجاح ے پرفوت ہونے یاصورت ش۱ اک گور تک میمراٹ بل 
قح نین ہرمقردن نکیا جاۓآ جار ے چلفوت ہون ےکی صورت بل میراٹ من حصہ ہے لیس میں الہ مدت 
ار تاد : : 
مام‌شنق۷ بھی قول ہے ۔ لام شانف رات ہی ںک اگ بورغ نت داش دالی حدیث اب بھی ہو جاے تے ھی جت 
دی بات مگ بکرم سے رد ہلا شال ےم رد ہ کرد زم مااہوں نے اپقول سے رھ اکریاظاور 
مور ہشت واش کی عد یت پگ لکرنے لئے تے۔(جائئ ترنزی: جلاول:حد دنم 1151) 











[ فیوضات رضویه (لرڈئ) 


شوہرا کرفوت ہوجا ےن لٹ ےکرد ول رکا 
(وَّمَنْسَمّی مَهْرَاعَشْرَََمَا َاۃ فَعليْه الْمُمَعٌی ان دَخَلَ بَا آز مات عَْقَا رن 
ِالحُخُزْلَِعَفَوتسِيم يد 7 بيَتاگُڈ الکن َبالْمَوٰتِ یھی الگا ح َء 
وَالسََیْءٴ تھا ٹرر راگ اک رر یع تو رون لها بل الدحُوِْ يها 
رَالْعَلرَوِلَي رٹ الْمَُّی) ِقزلہ تال ر ون حون قبل ا تمسُرْمنَّ 
ازۃ فیس مک کیہ تریٹ الززج البلت علی تن باخْتارہ وت عزۂ 
الْمَففُود عَهو اھ سِا لگ انز غ لہ ال ء وَشَرَط ان يَكُوْت قَبْالْعلوَةَ؛ 


21 کَالُحُرْلِ عِننَا لی مَا َنِنْ َء اللُتََالی 





رہہ 


ات بس جس ددم ما ال سےزیا دہ مقر رکر ےت شوہ بر ٹے شمدوم بر اداشگی لام ہوگیٴ .گال نے اس کحورت کے 
ساتدخو لک رکیا ہو یا ا ےٹچوڑ رک رفوت ہوجاۓ ١‏ ۔ائ کی تھیے: دخ لکی وج سے مبدل مو یر رخف ہو جات ہے اورمبرل 
گا ردگی سے بد کیا پردگی ش٦‏ کید پا و اتی ےادر(شھ ہر )سو تک و فا اف اتا کأَق جا< ےیل 
ھی تےا ہی انجا بک کرابت اور ککدہوچائی ہے ال لیے یلگا اہ ے تما تر اجک یت ثاہت ہوگا- 

اگ رشوہرنے وخول اورخلوت سے بیع کور تکوطلاقی دے دی ال گور تکو لے شد وہب کا نف حصہ لگا 1 ۔ا ںاد 022 
اللتھاٹ یکا فان ے: ”اور اگرقم ان کے ات محب تکر نے سے پیل ئل طلاقی دے دیتے و '۔ انس ارے میں تاس یل 
ا ھی طورپرتاریش بایاجاناے یکا ٹیس ایک عصورت ہہ ہے :ش9 جرنے اپنی ذ ا تکوحامل ہونے وا ی مکی تکواپنے ایا سے 
ساتحوفو تکردیا سے اوداس شی ل ایک پلو ہی ہے ذس کے ارے می عقدک یمیا تھاودا کی رف سال لوٹ آکی ال 
پارے میں لح کی طرف رجھ کیا جا ےگا ماود یی شرط ما نکگئی ے: : یطلاقی غخلوت سے پیل ہو جات چوک مارے 
زی لو بھی وخو لک مان ےج اک ہہ مخنقرجب میا نکر بی گےااگرالتنئی نے چا 


َيمَكُم إِ ال يِمَا تعمثوتبَصٍیرٌ(البقرہ>۲۳) 





تشریحات عدايه ( 





[ٍ فیرضات رضویه (طلام) (4۲ تشریحات سی 

اوگنم گودرتو ںکوان کے پاس جانے سے پیل طلاقی دے دیکن ہم رکر پچ ہو ہآ دا مہرد ینا ہوگاہاں اگ رت مب نی 
دی یام دن کے جوم عفرا (ا نات ) چھوڈدیں (اود دا ہرد دی ا نکواخقیار ہے ) اوداگ رم مردل یک ہی ان 
وڈ دوہ یرزگ دک بات ےاو۔ٗ پں میس بھلاک یکر غکوف امو شکرنا یوک کی کہ دا تھا رےس بکا مو ںکو دک 
داے۔ 7 
ال آ یت یں صاف دلاات ہے اس ام ےکر آ یت بیں ق عگود نکیل ہمت دکیامگیا تاد وصرف ددی کو رت یں 
جن کا کر ا لآ یت می تھ کیونہ ال لآ یت ی بین ہوا ےک دخول سے پل بی طلاقی دے دیگئی داد رگ رمقررمو چاو 
آ دھا مہرد ینا پڈےگا۔اگر یہا ںکھی اس کے سواکوئی اور تمہ واجپ ہوتا فو ووطرور وگ رگیا چاتا کیو ذو لآ و ںک دیتوں 
صورقل یش ایک کے بعدایک مان ہودجی ہیں وادل راز سے 
ول کیل ططا ق*کیصورت مم ضف مر تھا کا ھا تو 

اک اصورت مل جھ بیہاں مان ہودرتی ےآ د ھے مہ برعلا ءکاا ہماع سے کن تین کےنزر میک پپارا مہ راس وت واجب ہو 
جا ا پیخلوت ہویش میاں جو یئ یکی عاتم می مکان ٹن ہو ےد مبست کین ہوئی ہو 

امام شان یک پلاقول بی ہے ادرخاطاۓے راشدی کاخ ییحی می ہے بین امام شا کی روایت ےجرت این ع با 
ہے م روگ ےک ہا صورت بھی اصرف نصفہہممقررودی دیپ ےگاء امام شاف فرماتے ہیں می بھی یکہتا ہو اورظاہر 
الف کاب الل کےبھی بی ککتے ہیں_ 

ایا مل فر بات ہی کرای ردایت کے ایک دادیفیٹ بن الیل اکر چ رن پکڑے جانے کے تا یس این این الیظل 
سے ائن ال لکی بیاردایت مروگی ہے ٹس سے موم ہوا ےکآ پککافر مان می ہ>؛چرفرما تا ہ ےک اگ رورس خودالسی لت 
یں اپناآ دھامنگی خاونرگمجا فگرد بی تیاور بات ہے ال صصورت بی او رسپ معاف ہو یا ےگا ارک ن پان ف مات ہیں 
کٹ ہلوت اگ رانا تق چوڈد نار اے انار ے۔ بہت ٹف بن ای ای قول ے٠‏ 

مھ نکع بترن لککتے کرس سے مرادگودقو کا موا فک انیس بگمردو ںکا حا فکرنا ہے شی مرداپنا ھا حص 
جچھوڑ درےاور پچرا مہردے دےےجکن یق شا کوٹ اور س تو لک تقائکینئیس ء پھرف رما ہ ےگوہ ماف کر دے جس ہے ہاتھ 
رانا گر دہے۔ایک حد یٹ شی ےا ےورارنایدے_ 

ریت لی سے سوالی ہو اراس سے مرادکیاعورت کے اولیاء میں ہف مای ٹیل بلرائل سے مراداوند ہے۔ اورگی بہت سے 
مف رب نے یا عردکی ہے 

امام شال یکا جد یتو لبھی می جے۔ مامابویفہ وی ابی بچی نہب ہےءاس مل ےئا حکوباقی رکھنا و زد ینا وطیرہ 


یسب اون ےج اخقیاری ہاور ضط رد یکو کی طرف سے جم کاو ہےہ اس کے ما ییادے دنا چا یس ای طرح 
مد 















[ فیوضات رضویه ريم) تشریحات عدايه 1 
س کم رکے متا فکر دی کا شی ا یں 

۰ راقو ای بارےشں سوہ ےکساکی سے مراوثورت کے پاپ پھائی اوردولول ہج نکی اجازت خی گور تا اسر 
و ٰ 

ای مرا ہا کن +عطا ءا ئک مز ہرک وریہ زیدہن ضلم دا یمج کن مین ےگھی می مردئی ہک 
ان دووں ہز کو ںکا بھی ایک قول بھی ے۔ 

اام مل ککااددامام شا یکاقول یھی میا ہے؛ ا کا دلیل می ہےکدولی نے ہی اس تن کاحق را ےکیاتھا تاس جس 
تر فگرن ےکابھی اسے انقیار ہے بگواور ال کل ہی ریگ کر ن ےکا اخقیارنہ ہو ہگ ر مرف ماتے ہیا لتای نے موا فکرد ہے کی 
رخصت کور تکودئ اوراگرد یورگ دو کر ےقو ا کاو بھی معا فکرکتا سے ۔گرد گور تبفھرارہوہ 

حعفرت شر بھی بی فرماتے ہیں ئیکن جبٹأعی نے انیارکیاق آپ نے اس سے دجو عکرلیااورفربانے پگ ےکس سے 
ھرادخاوندی ہے کرد ہا بات پرمبا ہل ہکوتار چے تھے راتا تہاراخون معا فکرنا ہق گی سےزیاددقرجب ہے+ ال 
مےمرازکوریں دوفوں ھی ہیں فی دونوں ‏ سے اچھاددی ہے جوا ات وڈ رےہتقئورت انآ داع یھی اپنے خاو نر 
معافکردنافاونری اسے ججاۓ دھھ کے پچداہہردے دےآئی لک فضیلت نشی اسا نکو بھولوءاسے بارش گچھوڑ و 
کے شس وی ٠‏ ٰ 

این مردو پل ایک ردایت ٹیل ےک رسول ا لی اش علیہ یلم نے فرباالوگوں پرای کک ٹکھانے والاذ انآ ےگا وین 
بھی اپے اتھو ںکی چیزکرداننوں سےپگڑ لگا اورفضیات ورگ یکویول جا ۓےگا الاک ال تا کافرمان ہے اپتآ یں کے 
فف لکوٹنچولو: برے ہیں و ولوگ جو ایک ملما نکی خی اورٹگ دی کے وقت ال سے سیت دامو ا لکی چیزخر ید تے ہیں۔ 
الاک رسول ؛وڈیص٥ی‏ ا علیہ یلم نے اس مع ےشن فر ماد یاے۔ اکر تیرے پائس بھلائی ہو اپے بھا لی دہ ھلائی چا کی 
بلاکت بی حصہ رنہ نے ۔ ایک مسلمالن دو ر۔ ےمسلما نک بھائی ہے نار یچ نر اے بھلاکوں خروم ر تھے ضرے 
عون عدشیں با نکرتے جاتے ہیں ددتے جاتے یہا ں ککدداڑی سے میک ر ہے ادرف رات می ملدارو ںکیمحیت می بیھا 
اوددیھاکہہروفت ول مول ر ہا ےکیوککہ ج رش تی رای ککواپنے سے ایڑھےکپڑروں می ائیھی خوشبدئوں یس اوراھی سوارلوں 
مم دیکناء اسیو ںکیچفل میں می نے ہو راحت پا 

رب النا لین می فربا جا ہے ایک دوسر ےکی فلت فرامیش شرکر درس کے پا جب کہ یکوئی سا لآ ئے ونس کے پا 
دو وو کے ۓ خی رج یکردے۔ ١ر‏ تاگی شہہارے ا مال ےنیردار سے ءال پتہارےکامماو یراول پالنل 
اشن ہے ادا تیب وہ ہرایک عائ لکوال کک لکابدلردےگا- 


ے۔ 









[ فیرضات رضویه (ہلث) 
جب مرندہ ےکشر ملا مخ ہما یی . 
ال فان تَوَزَجَھَ ونم یمم لھا مھا از تَرَرَجَھَا لی ا لا مَھَرَ لھا قَلَه مَھَربطلَِ رن 
قَحَليهَ آڑ مات عَنْهَا وَقال می اجب شَیْء فی الَزتِ ء وَآکَْرَّممْ علی 
نَهُيَجبْ فی الأُحُزْلِ لے اق المَھرَ حلص حَقْھَا مک من تید ایڈاء کا تک 
ون اِسْفَاطه انْهَاء ون اھر وجوم عق السرُع عللی اکر وَالَمَا بر عَلَيَيِیْٰ 
حَالَة القَاءِ قَتَمْلِكَ اليْرَاءَ ذُرْیَ النقُي ً. 
تم 
ف لا گر مردنےعورت کے ساتھشاد یکا ادا کا مم نی ںکیام ا کے اھ شط اد ا اکور تکرش 
ےگا عورتکوررنشل ےک رر دا کے ساوح تک یت نی چا ےھ وزکفذت ہو ات ہے ۔ا ما نف راتے ںی * 
مو تک صصورت م لکوئی یز واج ب ٹنیس ہوگی چان ہے( شی شوانع میس سے )اک کے نزو یک دخ کیاعصورت میں نے 
(میشل )واج ب ہوتا ہے۔ ام شاف کی د یل یہ :مال طور کور ت ہکات ہے اوہ ال با تک صلاحیت ری ےک 
آخاز شا کان یکر ے ارد ا با تک صلاحی ت رگ ہےکدہآ خر اسےساتکردادرے۔ جماری لیے ے: 
شریت کےا کےاقبارےہہرداجب ہے اورا لک یاددقی بے ج ہم چپ ما نکر یگ یہ با کی حالت م کور ے۷ 
نا بن جانا دا وگورت محا کن ےک ما لک وی لیکن ال کاایارکرن ےک ما میس ہوگی۔ 
کے ذک ری صودر تن ام کانقی یان 
حفرتعدالہ من عق سے ردایت ہ ےک ضر ت عیدالل من سعود شی لن کے پا بھی سی ط رع کا ایک موا ہآیا 
یدرگ اقلا فکرتے رہ (اورسی فیملہ پیش ین ) اہی درم لکن مرتبہ اختلا فکیا( رت فور ہاگ رے 
بع) حف تی دای سودشی الم ےکا سال ہش میگ بیدا ےکر گور تکام جات ہہیا اکم 
کی ود ں کا داکرتا پے ضداسی ےک اور سال سے زیا دز بیگادت مرا ٹکیگھ ی سقن ہگ اورعر گج یگز ار ےکی اگ می ری 
راۓدرست ہاا کی رف سے ہے ادداگراس می بد ےکوئی ول چوک ہی از می ا ادرخیطا نک رف سے ے 
اشاددا ٣ار‏ لکل اشعلے؛آ لم ا خلانے ری ہں تہ اض سجسع کے لو ککھڑےہدے جن مہ جوا اور 
ابو فیا نبھی تھے رسب لوگ بو ٹے اےابن“ سعودچ مگواو ہیں کہ برو عبت داش کے مستاملہمیں رسول' سی لعل و زرولرنے 
اییای خر اتا یاکجم نے فیصلرکیا۔بروراعبت داش کےشو ہرک نام لال جن م رایت یراطع عق کت نی کال رین 
مسعودیی ا عنہی یک نکر خوش ہد ےکا نکافیصطہرسو یسل الشعلیہ ہل یلم کے فصلہ کے مطابق ہوگیا 
و وت 











:. فیوضات رضویه (طلامم) 
( ملح الودا ود : جلددوم :حد یٹلم 1) 
ححفرت عقبہجن ام شی الع سے روایت ہ ےک رسول یسل الش ید کے یٹس سے پو مھا ایال فلا ںکورت 
ے نیا حکر نے داش ہے؟ ای نےکہا ال رای ہوں پک رآ می ال علیہ دلہ یلم نے ایکعورت سے بیو مچھا کیا 
نلاںہئش ےئا مرن پر داش یے؟ این ےگہاہاں یش واصی ہوں اس کے بح دہ پل العلی دہ زلم نے دوفو ںکا فا 
کک ردیا۔پچلرال' نے ابی وی سے کب تک یکن ا لکا مب مقر تہکیاادر تا لکول زی دأنش چک عد یہی ش رک تھا 
اودا یکا جح تی ریش خاتاقاجب دہش مر لات ا ن ےکی اکرسولاذیسلی یہد لہ نیلم نے میرا یئ فلا ںعورت سے 
کیا الکن بیس نے نا لکام رمق ررکیااور ضرا کوک زی اب مت مکگواوت اک رکا ہو نکش نے ا کور تکوانادہتص 
دید یا ہے چوتییر سے لیے والا ہے چنا شیا ںکورت نے ا لکاد تصہ نےکر ایک اود ہم میں روش ت کیا۔ابودا و دکتے ہی ںک تا 
رن الخطاب ن ےآ خازحد یث ٹس اضا ہکا ےکہدسول س٥ل‏ الشعلی دآلہدملم نے فر مایا مت ری کا دہ ہے جآ سان جویزال 
کی روایت می لک رج لکی الال ہے رتسب سای ردایت بیا نک ابوداو کے ہی ںکہخا لباب ردای تی ہوک یکلہ 
۱ اس بات اس کے علادہ ہے ۔( من ابوداود: جلردوم :عد یش ہٰ۵۲٣)‏ 
علا یی ب یئز بد تی علیالرح کک ژں- 
اوراگرال نے میا می مب رکا کر ہی نہ بویا مہ رکش یکرد کہ بلام رما کیا تق نیا ہو جا ےگا او راگ رخلو جب ہوگئی 
یاددخوں ےکوی مرکا ن2 رش واججب ہے بشرطیکہ بعدحقدۃ پیش می لکوگی رت نہ پا گیا ہواوراگر لے ہو کات وعی ےشدہ ہے۔ 
بٹی اگ رقاضی نے مق کرد با تونق رک داد ہے اوران دوفو صوراں می مرش چتیز سے م کد ہوا مکی جا ۓگا- 
اور کرد ہوا پگ خلوے“ تھے ےط موک ان روثوں صوروؤں' میس بھی ایک جوڑ کیٹا اواجب ےق اکن پاجاہہ 
دو پا سکی قبت تصفہرنشل سے زیادونہ ہواورزیادہ ہو ہش لکانصف دیا جا اگرشو ہرمالمدار ہواورایا جو ابھی شہوجھ 
دم ےم قب تکاہداگرشھ برفتاج ہواگ رم دوگورت ووول مالدارہو ں2 چھڑ ای در کا ہواورووفو لتتا رح ہو لو “مو لی اور 
ایک مالدارہ ای کیتاع قدرما ید (جھ ہریرہ غاب الا :با برع ٣بگل:عاءرقاعیلاہور)‏ 
دوگ سے پیل طلا تی دینے میں سامان دی ےکامائن 
نز مت بل الدحْْلِيَ لها لسْهَة رام تعالی وه علی اریيج 
تزۂ چر۱ لاثم ذو الممَةرَاجبَة روَا لی الامر زونہ علدث عیب ۔ 
رم 
یز تخل ے پیل طلاقی دے دیتا کے ری صورت می کور تکو مال ومتاح دے دیا جا ےگا ا کی دلحل 


سےے۔۔نلٹ۔ مم 

















فیوضات رضویه (مغم) 
اتحای کیپ بان ہے تم ایس دسا وسا ماع دے دوصاحب یی نت پا ا کی حقیت کے مطاق لام ہھگا'۔ بی یں 
ساسا گیا شی اجب ہو کرام کے میگ طرف رر کیاباے ھ اماک یلین اتا کاب 
شل از وخول طلا قکیصورت می کورتوں براحسا نکایان 
لماع لیم بن کن تا ماق ت 
لی الْمزْیع قَدرُہ رَعَلی الْمْفیْرِ فَتزہ تََا با 
۔(البقرہہ )۲۳٢‏ 
تم یو مطال یں اگ وو لاق دوج بک کت نے ایک ات ن لاہ یاکوئی مب رمق رک رلیاہواورا نک یبر ےکر 
دو ۔مقدود وانے پاش کے لال اورشدست پر اس کے لی صب وو رھ بر ت ےکی چز ی واجب ہے بلائی والیں پ 
(کنزالابھان) 
دفوف یکل طلاقی دۓ ہر رش اتی غراہب 
حافظا مادالد بن شال ھت ہیں ۔اےامیان والت جب ایھان ول عورت سے ڈیا کراو ریس بات لکانے سے پی کی 
طلاقی دے دوقان تہارک طرف سےگوئی عد یش جوعدت دوز ار تم ہیں 027 


رو 


۶ یضة وَمتدو وق 


سُا لو فَریْضَة و 
رُوْفِ کے 








سعیرین می بکاقّل ہ ےک ود ازا بکیا یآ یت سور ۃیقر ہک یآ یت سےمضسوغ ہو سے ۔قعفری یکل بن سعراور 
ائواسیدرفر مات ہیں کہ وسول الڈص٥لی‏ العل پیم نے رت امیہ بشت ترفیل سے :کا ں کیا جب دہ رخصت ہو رآ می اورآپ 
نے اپنااتھ بڑھا یا گویااکی نے براما نا ہآ پ صلی الیل علیہ وم نے الواسید ےفر ایااے دورگی ںکڑڑ ند ےگروشحصتگرو 

تیراتول یہ ےکیصرف ای صورت یس مو اد کے اسباب دمتاںکاد ینا ضردرری ہے گور ت کا وداج نہ ہوٹی واور 
یھی مقر ہواہواوراگروشول ہ گیا ہوق مہ رشل نشی خانران کے سور کے مطابی یناپ ےگا اگ رمقردنہہواہواوراگرمقررہو پکا 
ہواوررقصت سے پیل طلا قی دے دےا ہآ دھامرد یناپ ےکگااوراگ رصن بھی ہوچگی ےت را مہرد یناپ ےگااو ری تن کا عون 
ہھگا۔ ال ال مصیبت ز دوگور کیل تہ ےننس سے نہملاپ ہوانہ متمردہوااورطلا قل٣ئ-‏ 

رت اکن گمراو رجا کا ول ے کت علا وا یکو سب جا تے می ںہ پرطااقی والعور تک دن ود ےد ینا پا 
اان کےسواجومب مقر کۓ ہو ۓے نہوں اورن نماوند بیوبیکایل ہواہوہ کچی مطلب سور۳ از ا بک ال ںآ یت خی رکاہے جواسی سے 
پیا یآ ی تکاتی رٹ جیان وی ہےاورای لج یہاں اس ام صور تکیلیافر با گیا ہ ےکسا می رای دسمت کے مطا تی دی 
اورفر یب اتی طات کےمطااق- 

چڑتھت ھا تم 











[ فیوضات رضویه (مائم) 

تی سے سال وا ہ ےک یراسباب ندد ہین وال اک یاگ رف کیا جا ۓےگا؟ ق٣‏ ےو 
رےدے :لاق ال بارے مم کور ار کاگیاگر ےواج ب1 2ق نوک ن دای یتر لن 

امام امکامسلک ہ ےک ہب مکیامطلقہ کے لئے یق ہے اور یہ ہرایک کے لع واجب سے بی ول حضر تی شی انذرعند 
سن بھ کی سعید من تیر ابوا بز ہرک رت ال علیہ وخی رکا ےا نکی نل یآ یت ہے : 

وَلِْمُلُتِ تَا بِالْمَمْرُوفن كٌَ لی میں0 ا قرآن+(241:.7 : 2 

ول ق الکو منا سب رٹ ےر چد ا جائے یہ پرزگاروں داب ے٥‏ 

ھا لی قُلْ لزْوَاجِك إِن کلم ترذی. العیٰۃ الد و یھ الین امتعَکن ر 

اسشرزخگن سَرَاحًا جَمِيٌلا .زالاحزابء۲۸) . 

اےغیب بانے والے(نی) اپ یپیوں سے نریادےاکرقم دنا کی زندگی اورا کی رئش جا ہتی جو ,1م ں میں 
مال دوں اورائھ یر ٹھوڑروں-۔ 

جںعورت کےساتحد بعد لیا دخول پا خلوتسجہہوئی ا سکوطلاقی دک جائے و یسا مان د امسحجب ہے اوردوسا ما نتلن 
کرو ں کا جوڈاہوتا ہے یہاں مال سے دی مراوے۔ جم کور تام رمقرر نہک گیا ہوا کال دخول طلاقی دکی تو جوڈادینا 
واجپ ہے۔( نز اک العرنان:ا7اب:۷۸) : 

اسلام نے عور تکو یقن دیا ہ ےک طلاقی کے ببعردہ جس بتک ععرت میک ے٠‏ سی سرت 
تک سے میرالٹث گی :ین ط رم خی رمطلقہ ید یکواتی ہے- 

ماما نال وقنۃ عفر مات می سک جب کگ اک نے شمادی نکی ہوم حرت کے بحدیی میراٹ می حصہ ےگا ۔ی 
تقو لک می بر ےکی ھردی ہےہ او دا ٹل بینگا کہ چا سے ا لک طلاقی د نے وت شھ ہر ینار ہو ان بد دو ال سل ےکش ہرک 
اٹھی اس روک ےکا اور رجر ےا کے اق ا تا ہاور ا کمن ے :وا اہ ںک وج دگی کے نقیراودبلای ۱ے 
نبہرےء ×٠‏ 
نول ے لے طاا ژ یدۓ تعابط افق 

ا انی رعش کے یی :اعم اس بیتفق ہی ںک جس عورت سے دخول نک امیا ہداس یک طلاق دی 

سے ای طلاقی پائن جو ای ہے:ادرطلاق د بے دانےکواسی سے جو کا حاصل نیس ؛ اس ےکر جن عر تم لکیاجا کا 
ہےاوردخولل تق لکوکی عدرت" 72 ای : 

اس لی کاو بحاندوتھا یکافرمان ہے :اےایران والو جب تم مو کورتوں سے کا حکراو پچ ریس دخول ےچ طلاقی 





ض3 رے_۔۔ے_۔ ےہ ہے ت ےھ _ کچھ تھے ہس ےا 















فیرضات رضویه (جلرشم) 
دےدوٹھتہارے لان پرکئی عدرتنیٹش ے دوعرت ارک میں لاب( خر ۲)7 
کی ا گآ پکاسابق فاونرآپ سے رجو ےکر چا ال کے ما تصرف ملا ایک ہ ےکمدہآپ کے تر ۓ 
بہرکےساتھ انا ٤ر‏ لے 
ملق خلوت ہد نے کے بعدمپردی میں برا ہب ار اعد 
چپ کے پا بی ہ ےک کال مب رداجب ہوجا ا ہہ چنا وی نےگھی اپ یو ےج خلو کرک ہیی دوافی سی ہے 
ائچد نے یااتیاکرنے والے یچ کے ایرصرف دونوں می خلوز ےک رلیس او کور لاق ہوجا ےتا سے پودا ہرد دا مگ 
اکن را مد عم ال رکچ یں :تل برکہ جب مرداتی مدکی ےک عقدثاع کے بت رخلو تک نے لا کا '؛ردیناہوگااورور 
عدرتگگی پور یکر با اہ اکرانے ا ے جا نی کیا ہو: خلا وراشد با سے بھی مدکی ہے۔ 
امام اہ اوداشرم نے ذدار ئن اوٹی سے روای کیا ےک :خلا داش نے پیم لمکیا :جن نے درواز وب دکرلیااردہ 
مگ اکر ندد ایق اس پز ورام رداجب ہوگاءاورعر تھی واجب ہوگی۔ 
اوراشم نے اضف سے بیاگی روا ت کیا ےکہ زعمرادری اورسعی من مب اور زی ین خابت سب کے پا کیرحت 
بی اوراے پودامہردیا جائیگاءاوربیمعاملہ جات مشپور ہیں اوران میس ان کے دو ری کسی ن ےی مخالف نمی ںک تو اس ریہ 
اما برا۔ ا(7 رر وو : 
ام اترم الف سے ایک ردایت کرک جا ہے ج ایک قاعدہاوراصول ہو چاہے دہ کے یں: کال نےعورت 
سے دہ می وعلا لکرلیا وی اور کے ییےعلال :تھا :اس لیے ان ناہے :اگمرمردنے ال کوشھوت کے سا تھچ وا یا )کاکوئی حد 
ون کے عاداکو اور دا ملاش مگ ددئودت پورےہہرکی تن ہوگی یوک ائرنے دویھعا لکرلیاجواس سےعلادہ 
کیا اود کے لیے علال ینس تا۔ 
ای :ا پر اکر پ نے بیوکاے وہ امہ حا لکرل یا اس کے لے دامہرداجب ہوگاء اور ںکرعدر تھی پل 
کنا ہوگی. ّ 
دوم: مطلق کور ت کن ما امک ہےک رد واگر باغ او ند ہو2 اپ مر ٹیس سے چو تص معا فکردے ٦‏ کن الات وتوا کا 
فرمان ہے :گر یکہ ہما فگردیی. ‏ اودابی رح جس کے اتھیں نا کرد د ہی بی رع موا فکرسکساے ماس 
ٹ اختاف ‏ ےک کیا اس ے مراد اون ہے اکور تکاولی؟ 
اویفہاو را حدادرشانتی کے نول مس اس سے خاوندمراد ہے چنا چا ےت عا ال وش فبرعا فکردےاور ٠‏ 
اے مطلقکودرے کے یھو رے. 
ادرامام ما تک اورامام شاذقی می رقول میں اس سے ول مراد مم ہیں چنا چا قحال ہکس اتی ولایت کور کا 
پت بد 












فیوضات رضویە (ملمم) 
زرفم جچوڑکاے۔ 
این رام درا کے یں :الیعلمکاا لاف جےکرواع گوس کے پاتمیس امام اکا اج رخہب بی ہےکہ 
ہس سے مراد ماود ہے اورامام ما نک اودیگی اوران عباس ریش اڈ عن ےکی بجی مردکی ہے .. کیوک ہاش یز دی ل کا فرمان ہے: 
باود بک ما فک دوبیآئ اک زیاددقریب ے *اورودمعائی جوا بی کے زیادوقرجب سے دو مماوندا ناف محا کر دےء 
رب یک ولاودتکامال متا فکردے لق کے زیاددقر یس ءاوداس ےگ کہ رق یو کامالی ہے ءا ےد ج لے 
ہہکرنے اودشہ یا ماف فکمرنے کا مالک ہے بش طر عور تکا دوسا مال اورال کےتوق موافنجی سکرسکتاء اور ای طرح 
مار ےد بھی .(امنقی ان تام( ۹1( 195) 
ما عور تکا نی انم 
ووالمةَُ وپ تن كرَِ یك4 می دز رَعتَار زَبلَعنَة رَهڈ ابیز 
مَرٰوِیٌ عَنْعَانشَة وَابْنِ بَا رَضِی اللّهُعَنهُمَا ۔(اوَقزلة من کلوَۃ یق يِفَارَڈِلی 
اَبْتکَر عَاليَ رَمْرَتَرْلُ الْگریِي فی الْمَة وَج لباق َكمٌ تر الین 
وَالصٌحِیٔح آنه آنَه یر َال عَعََايالَس رَهُوَقَوْله تَعَالی طعَلی الْزیع قَدَرُۂ وَعَلَی 
الْمفْیرٍ قَترٰه بر تھی لَ مرا ذ عَلی ضف مَھُر بئْلِهَا َلَأتلقُص عَنْ حَمْسَے کرَاهمء 
وَبُعْرَف ذِلِكَ فی ا 
ہر 
تچ یہاں اتال ہو نیوالے لفظ سازوسا مان سے مرادل ال کے تی نکپڑرے ہیں کرت او ھن اور چادر( تی تہبند )تقر 
موم سید د ھا تکشصد یق ۷۷ او رتحضرت این عبال ۷ کے جوانے سےمتقولی ہے۔ مصنف (امام قد تین ھجھی ‏ یکہا ہے :د٤‏ اس 
کی مائنلرلباس ہوا میں اس با تکی طرف اشار ٥کیا‏ گیا ہے ال با ے میں ور تکی عال تکا انبا رکیا جا ۓگا'اور وجب . 
اڈوس مان کے بارے یی اما مکرٹ یک بھی بجی رائے ہے کیک ینگ کےقائم مقام سے را :ای بارے ملمرد 
گی حا تکااتقبارکیا ا ےگا کڑس ک ےم پل ہو کے اورووا رتا یکاریفر مان ہے : صا ہب حیشی ٹل برا کی حییٹ 
کے مطابق اور ہل برا سک حقیت کمطاق' ' ربیل شتفیاسمازوسامان )ا لکورت کے مبرشل کے نصف ےزیاد گال 
اور یہ چان ددجم ےکڑڑیس ہوگا وریہ بات ہے ا٥ل‏ “نشی امو یش جائی جا گے 


27 
() اخخرجے البیھقمی فی ”السٹن الکبری“عن این عیاس رضی الله عتھما' واما حدیث عائشة لم یجدہ مخر جوا ”الھدایة“ انظر 





سے___ ۳ ۲ ۲ 











فیورضات رضویه (م) ا 


”الدرایة“ )۲(٦٦/٣‏ الآیة رقم ۲۳٢‏ من سور البقرۃ 
جحفرر تا بن ماد سے روایت ہے کرای کآ دی نے پارگادرساللت ما ب مل ال علیہ دا لہ عمش اکرش کیا :گور 
کا اون رک یا ہے؟ 7آ پیل اف علیہ ال ہولم نے فر مایا :جب تودکھا ےتا ےبھ یکا ئۓ ء جب خود پا ےنگ پناۓ, 
ای کے مضہ پزضہمارے,أسے بران اورک کے علا ایل نکھوڑے۔ل این ماج تاب الگا ) 
علامدھلا الد یکا سای تی علیہ ال رح گت ژں- 
ادراگ رق داجب ہوا آ پیا علیۃآل یلم ا اسفیا نکی اجازت کے اخ ال نکی اجازت رات سم 
فقہاء نے عورت کے ا لت نکو زصر فق رہن وسنت بلمہاجماغ وی طور ری خاب تق اد دیا ۔ الا سالی کے مطابتی :ہا تک 
ابا سے دجو نفک مالمہ ہا ال سکس یش پور امت کاابمار ےک خاوند پ ید یکا نققہواجب ہے ڑطور شب یر 
بد یکا نحقہواہجب ہو نا اط رہ کردہ زاود کن کےعطود پرا کی قیدنکا ٹل ہے۔دوسرے کہا لک قیر کا کان ھی 
اود یکولوٹر ا ہی اہفراا لکیذال بھی اون کے ذ می ہوٹی جچاچئے ا اکر پک کفال کی ذ مردارگی ماود پرنڈالی جاے 
اورضرد وخ فو کا کے باعث پا پگ لکیکا از ال ضر وو اک ہوجاے“ ٤گ‏ ہا کا ویو 
وج ےک ہاش یکا خر چرسلانوں ے متا مال سے مقم کیا گیا ےکبوکہ دہ اٹ کےکام می یھو (ردکاگیا) اہی 
دوم۔ ےذ زی ےک ای کرسکنا ای کاخ جات ان کے مال شی ءی مال سے جع بے جا یں گے۔ اط رر یاں 
(عورت کے افقریں) ہے۔( کاسالی ‏ بدائع فصن تع .8ھ : 4)“ 
میاں یوک یکا بر ری حون مقدارپرداضشی ہہونےکابیان 
اتوھ زع وس لھا مایا علی تبیہ لها ِنْ دَحَل بِھَا اَوْمَاتَ 
عَنْها ء وَانْ طَلَققَ بْلَ وك تل لع وَعَلی قَولِ اَی يُْسُف الو ِضٹ 
ا الْمَفْرُوضِ رَهْرَفَوْلُ الشَاِیي :اکر و فَيتتَصَفُ ال کت 2 هذَا 
رض تین للوَا جب عق وَمُو مر الٰممٰلِ وَدكِكَ ا بَعصّفُ گذا مَا َو مَْر مََرِلتةُ 
0رر یی راد زی سرخان 


جت انف سک یعورت کےسا تجحد شاو کر نے اوداس کے لے پر ن ہکم ے او پچ ردووں پا 2 ایک داد 
راشی ہوپا میں دو مقدارکور کو گی اگرمردنے ای کے سامح کرک اوراےپچھوکرقوت ہوگیالکن اگ مردنے ال 
کے ساتححب تک رنے سے پیل اے طلاقی دے دئیتذ ا گور تکوساز دسا مان ےگا 


ا 











فیرضات رضویه (ملاػم) (ہ4>۳ 
امام ابو یف کول کے مطابنی اسے اس نے شد ومقرارکانصف لگ دہ ہیں۔ ا کی 

وج ہوے: ذ نقدار ٹی شدہ نف کے ٹیل کےمطاقی ا سکاصف اداکیا جا ےگ ۔ ہوادئی ول بے :یفن (نےشہ 
مقرار )ال واج بل“ شی نک نے کے لے ہے جولقرکے تی میں ہوا سے اوردہ من سے اوردو ضف نیس با" جوا کے 
مر دعقام یب ہوا( لکائھی بج یم ہوگا) ابو نے جوا تاد کی اس سے مرادیے ہے قد جھ چیزفرش ہوئی ے 
کینل دی فرش تارف ے۔ 

شر 

رہ می مفردبدجانے کے بددت اہے ور تا نکواتھوڑے سے یکرچوڈدےصافکردےای سے دست بردار 
بوجا ٤ف‏ مال جیدگی یش ے کا کو گنا اویل ہطحخرت جعفرئیف ماتے ہو ںکر لوگ اق ارد تے ہیں پرنکن ہےکہگی ہو چا ےت 
اکرورت اپنا فی تچوڈ در ےا جا ہے :امام اکن جرہیی او لکوپپن کر تے ہیں برت اکن عبائ فرماتے ہیں ھرادیہ ےکر 
کی مدکی ود اس کےجو ان ےکردےپلراسے مان اورا نگ بون ےکا پداہودااغتیاردے لرارشادہوتا ےک راد یلیم کیم ہے 
ان کا خکام یش جوحعلت وقرمت کےیتعلقی ہیں جو تی ہیں اور سکتیں ہیں 
آخار کے مطابق وفات نماوند سے سو طہ رکا یان 
حعقرت نان سے ردایت ہےکریمید ال اناگ رک نک ماں ذید جن خطا بکی ای عبداللرم نگ رکے بی کنیا 
ہیسآ کی دوم رگ ےنگ رانہوں نے اس سےعحب تی لکی شرا نکا مب رمتررہوا تھا قذا نکی مال نے مہ ینگ عخبداللہن مرن ےکہاکہ اب رکا 
ا نکواہخفقا نیس اگ ہوتا ہم رکون سے رش کر تے ال نکی ماں نے نما تاذ یکن خایمت کے سکیل پر رکھاز ید نے ہفیصلہک اکا نکو 


مڑکیں ےگا لت ہک سلگا۔ 
عفر تکرب نعبدالعزیز نے اپے عائ لوھک ہہیا کرد والا باپہہویاکوکی ادراگر خاوند سے پچھوقہ اہ یہ لم هک شرط 
رذ دوکور تکو لگا ارطلبکرے۔ 


رت امام ما لیک ٹ کہ اک ہنم کور تکا ا با پکردمے او دای کے مہر* 2 ا کش رمکرے اگ دوج رط ای ہویم 
ےکی میں یا ہد اتد ضباا سک جن یکو ےگا اگرچاے۔ 
تراما ماک ےک یٹس دی :ای۷ نیا حکرےاورائ ڑ کےکاکوگی ذ ای مال ضہہوق مب رای کے باپ پہ 
واجحب ہوگااوراگرائ لڑ کےکاذ اق ال وق اس کے مال می سے ولا یا ا ےا نگ جس صورت شی پا پکبرکو اہن ذ نےکر نے اور 
یا کی پلازمہگا جب دہناپا ری ہواورا پے یا پک ولا یت میں ہو۔ 
حضرت امام ما لک ےہاک می رے ناد یک رع دینار ےکم می ہوکمااو شرع دینارگی چو رک ملزا ات ھکا ٹا جا ےگا- 
(موطاایام الک : جلداول :حد یل 988) 











فیرضات رضویه (لنم) ‏ (×ی 

رکےع مک کے باوج داندقا دا ےکاگم 

عطامسائ را عکی رجم ران رت ہیں .:اگرم کا نام نلیا جا ےفعا ماب چیم کے ہا دا جا ہگ ا کی لیے 
کرای زدی لکافربان سےاگ رق عورتقو ںکوییپتھللاے او ریب مقر سے طلاقی دے دوقبھ یتم کو یکنا کل ءہاں ایپ 
نہ یھنا اکرورو-(الترە, 236) ۱ 

اورروای گیا چاتا جےکراین مسجودریشی ارت نما ے ایک ا ریش کےیمتحلق وریاط تکیا مس نے ایک کورت ے 
غاری ای ادا کا نر ٹکیا ایا اور شربی ا لگورت سے دخو لکیاا ورای حالت می فو گی تذ این مس توورتی ارتا یئنہمانۓے 
فرایا :1 ا ود تک کلل جقامر جانا منزق اس ےک اورندئی زیادہاودالگورت پرعدرت ہلوگی اور سے وراش گی 
کلگی مقل بن سان ھی شیا تھال حا او رکٹ گے رسو لکرمیصسلی ایشیلم نے بروں ہنت داش ظرماریگرڑں 
ٹیس ےکی کے تلق پالئل ددی فی کیا جآ پنےکیاے 'اسے ابودادداورتخرگیانے روا تکیا ارت فدکی نے ا ےک تر قراردیا 
ے۔( می ان قرابہ ٤رح‏ ےک۱۸۲۷ بردت ) 

پیم رکے نیا عکو ا تی کایام دا اما ہےءاورا کی د شی ہیں 

بپ تم : تقولیضس بضع : کویٹس ابی بی یبر حکردے؛اور کہ :نے تیرےساتھ انیٹ کیا شاد یکر 
دی اوریظاطب کے :می نے قو لک رک ءاوداس ش ل ہہ رکا کر ہکیاجاے جی اک پ کے ساتھہواہے- 

دور ام : تفلی الہ :یک رحقد میا ہم کا ذکر کیاگیاہولنکن ا لک تین او رق یدنہ ہوک ہوکیکتنا دا جاڑگامٹزا 
ددلہاد یکو کرش قا راد رثا متام پا اہو گے یا چلردی دواہاکو سے تق آپ چا ہی مہراداکردبیں یا ال ط رح کے اور 
الا ان دوفو ں صودتاں میں م یرش دیا جائیگا۔اودہ شف لک یت یرقاض کر بیج ا لاف اوخزا ام ہو دو اگردوقاضی کے پا 


۱ جا لقیر تق کسی برای ہو جا“ یس ت2 بھ یکو صر جع نہیں نی لن دوفو کا ےکی اورکائں_ 


تنولیضس اغح 3 ےج او رف نی الم رک بھی ہے ال عدورت می کور کو حقد زاب می کہ رن س ےگا ء او ا کو حا اکم اور 
ای تو نکر کے لاگوکر کا ذو اگمروو ایس سے پ ہی دوفول داصی و جانمی تو جائڑے۔ 


عق کے بعدمپ رکےزیاددکر نےکامیان ۔ 


مال طإَاِن زا5 ليَا فی الْمَھْرِ بَمة اَی لرِننۂ الرٍ5ڈً4 لا ِزكرَء وَسَتَڈگُرائی_ 
زِيَاقِ الم وَالْمْتمَيي ان کَ الله تَعَالٰی ت اذا صیَعَت الريََةُ وط بالات 
بل الذَُزلِ) وَعَلی قَوْلِ اَبىْ يُْسْفت اولا تتتَصِفُ مع اَصْلِ ایق عِنْتَمُمَا 
َخْتص بالْمَفرُوضِ فی الْعَقدِ وَعِنَكة المَفروض َعدَه كالمَفرُوض فیْہ لی مَامَرَٗ 


سو 











ڑممہ : 

فرمیازاودراگ قد ہو چانے کے بعد ذعورت کم یش اضاقءکرد ےو اضانی اداشگی اس پر لام ہوگی اس بارے شل 
با زفرکی را لف ہے۔مخنقری بگراولتھالی نے پچ ا رشن اوررشن ]شی دہج جو قبت ہواورو: زج کی قبت د اگ 
ہو )ں اضا ہن ےکا پٹ مل ال ت اذ رکر یں گے اور جب پیزیاوتی درست ہوگی و دخول سے ید کی طلا کی جرےےے 
ساط و جا ۓےگساماابولیصف کے پل قول کےمطابق ینف ہوگی جیا اصل ہرہش ہوتاہے۔ ا کا وجریہ ہے :ان 
:دوفو عظرات ]شی امام اب وحفیفہاورابا عم کے نز یک ) ینصف اداشکی عق می لے شمدومقدار کے ساتمشن ہے جیا نام 
ابوپسف کے نزو یک قد کے بے شدہہونے دای دارم یش نے شدہمقدارکی مانند ہیا جی اکہیہ بات پ یز ری 


ٍ۹ 0 اعدم ضرورت 
لام خلا الج ضف عل ال ہلص ہیں ۔اوداگرمبرمق بد تاور بعدرہ شوہ اس کے ولینے جو مقرار بڑجھادیی بل 
پنقدارنیشے ہر پر واجب ہوگئی شر کہا یکس می عورت نے یا :لغ ہو۔قوااس کے ول نے قب لک لی ہواورزیادلی گا مقدار 
معلومہواوراگرزیادتی کی مقدارین نکی ہو یس :شاک نے تیرےہہرم زیاد ٰکردیی ہے اودیر نہ جا کے٠‏ 
سے ہوے کے نیےکواہو ںکیبھی عاجج نیس ہال اکرش ہرا نیا کے وت کے لم ےگواہ درکار ہوں کے اگرعورت 
نے ہہرمحا فکردیاباہیرکگردیاہے جب گی زیادلی وق ہے۔(درغتار تاب النگا اباب مہ رن ”ا طل۰٢۳2٣ءنیروت‏ ) 
گور کے کے ہا تےکامعاف بدا 
روَان عَطّث عَلهيِن مَهرفَامَم الع ؛لَكٌ الْمَه>ْرَبَقَاء'حَقْھَا وَالَْط بُلاقۓ عَالَةً 
اق“ 


رم : ۰ 
اگروزت مراکوا پت مرکا نحص ما فکرد ہق اق یر کنا درست ہوک لک وی یہ ہے زع گور ت کا ہاو ریگ 
بقا کی حالت یس م لات ہوئی ہے 

شر : 

ال اع یی ےکہہہردعی زاداکیا جا ےکی جاک نے بیو یکہاتھا بن گر خاوندادر یدئی دوٹوں اس ک خلا ف یھر 
اس مکی از یادقی تق ہو جا یق ای اکر نا بھی جانئے۔ .- 

ان یچےکرابتال یکا فر مان ہے :( اود مقر ہو جانے کے بحدقم آ لی لکی رضامندکی سے جو بےکرلواس میقم پرکوئی 

















[یعاترح رت جب 
گاہس )امام( 24 ) ۱ ۱ 

ا تھی راو تھالی ا کی رم کے ہیں یا ہک کی :اود ادلی جش ضا مندکی کے ساتھ ای اکنا چائز لم 
مقردہہ چکاہد۔ تی ال یھی رج دش ۲۳۵ وررت) 
+تزوہلضورت یس ات خاش ک ےو یک اکمال رکا / 

علامسائ قد ام وی رس ال کی ہیں۔ جب ماوظاپ پا کپز وی ہت لاق خاوپرعدداجب بوگی اود کرزامن 
انم با جائنااددائ لک یکاہ جو لیس ہوگی,الا یرکہدہا تہ ت یکو نل پیٹ کرے با حا نکرے :ا وراگرودیا رگزا یی 
نی کرتا چنا نکرنے نشی ہیں اٹھانے بھی از ارتا ےت ایپ بیسب لازم او لاگوہدگا نام مالک اوراام شی 
مال رکا ول ے۔ ۱ 

ا کی ریکل ال جانہ تھا یکا یف مان ے :او -لوگ کال نئودقں پرذ ا کھت گا یں پھر چارکوا ین دک نگ 
ای ایکیڑے ئا وا دی ان یگوہ یچیقول کرد ینان ئگ ہیں(الئر(.(۸ ٠.)‏ 

اور یگ فاونی دورے کے یے ام ےہ فا ونکوائں لیے خائ ٹکیا ےکرائلکانعا نکرنا ]سس اھ گواجی سے 
ان مقام ‏ کلعانکرنے سے اس بعد ایی ہوک اودد:فا ترارش دیا جاور ںکیگوائی رڈ ہوگی۔ 

اوراں ل ےکی کسی ای ماف مان ہے۔ نل بی کر ووگ رن پکوغد گی 'اور جب انہول نےلعا نکپاتز 
آپے نایا :دنا کاعطاب؟ فرت کے عذاب سےآ مان ے 'اورا ل ےگ ک ررقت لانے والااپے پل 
سای پرفدلازم لس چتاچ دب دوش روغ دی پیٹ نکر ے3 جکال را پعدلا نماد 

(أخى ئ٥‏ -میرت) 

خلو تک ہی صورت ٹیس مہرکامیان 

( وذ خَلا الرَجْل بائرایہ َََس مھ تارع بن الْرَطو تم طلَّهَ َليَ كَمَال ال 

َال النَِفی لا شف المَھر :و المنئرۃ عَلِْ لم یز مُسعوی بالْوَطء فا 

ّدر ذزتۂ رت اه مل کل عیٔٹ رلنٹ ری رك زنلى 

اگ علي فی اي افیاز باج - 
رم 
اورپ شھ نیدی کےم اوخ تکر نے ظر کرد پا لمح تکرنے می کی چز رکااٹ ظہ گرا کے بعد ووگورتے 
کوطلاقی دی ےت اب ا ور تکوپہدا ہر لےگا۔ بی حر ت امام شانی رم نے فر مایا زا ور تکوصف مر لگا ای 


کت کی 








کی وہہ ہے :ڑا کے ذد لی نے شد :او حا فی لک یاگیااس لے اس کے قیم ہرم کزنیس ہوگا۔ جار دشگل ىہ سے عورت 
نے بل( شی بضع مرد کے پیر دکیا کوک رکاو ٹف تی اور اس کورت کے اس یس اسنا تی قااس لے اس پدل ( یق ضف کی 
بجر سے ائمائور ت کات پقنہہوجا ۓےگا'اورائ توق کیا جا ۓےگاسودے پہ- ۱ 
2 
حر تسم رین سیب سےدوابیت ہ ےک تعفر تم بن خطاب زشھی ا رعن نے مکی اکر جب کول لٗ ںیئ ے ےنا 
کے اورلو تھہہو جا ےت مب رداجب ہوگیا۔لموطا امام مالک :جلداول : حد یی م: 989) 
علام عل الین تی علی ال رح پگھتا ہژں- 
زٹی یاخلوت مجح یاددفوں میں ےی یا موت ان سب سے ہبرم دک دہو جانا ےکہجہہر۔ ےاب ال می گنیس ہیی۔ 
پنیا گور تکوطلاق بای دی اور عوۃت کے اندراس سے پیا حکرلیا یع ریخیردخول دخ رہ کم کد ہو جایگا ہا گر 
صساح بت نےکل باجزمحا فکرد یا ماف ہوجائۓےگااوراگرب رح دنہ ہواتھااورش ہرنے طلاقی دے دی نصف اجب ؛دگا 
او راگرطلاقی سے پیل ہدام راداکر کاو ضصف از عورتکاہ وی اورضف شو ہدیس ٹےگاگ را کی دای میں شرڈبی ےکلہ 
. پاعورت ای خوٹی سےپھیردے پا قاضی نے دای اعم دے دیاہواورہرددفوں ہاش نول شوہکاکوئی تصرف اس میں ناف نہ 
ہرگ ملا ا ںکوپنءہیرکرنایاصد کرنا چا انی سکرکھا۔(ررفتا رن ٣گ۲۲۷ءیرمت‏ ) 
اتا فی رٹل ہہ ہے :ظورت نے ا رکابرل(معنی بضع ہ مل طور رد کے پر کرد یا ا رر ےلدریان 
یکو رکاو ٹن ری ارت اگل می اتنا بی تاس لیے دی میں ا عور ت کاخ م وک دہو جا ےگا ہنس طرع 
خر یروف یشت یس ہوتا سے فوخ تکرنے ولاف وشت شد دز جب خر بدا ک جوا ےکردے اور قش لیے شش 
کو رکاوٹ نہذ خر یدار یق تک اداشگی ازم ہوچائی ےت ج سر فروخت شد تکاس ردکرن قب تک ادا مگ کو 
لا مکرد تا ہے۔ ایر رح یا فی س بھی خلو تمہ رک ادا ا یکولاز مک رد ےگا اوراں خلوت کے بعدراگرشو ہرطلاقی دے 
دا ال کے پورےہ ہرک اداشگ ازم ہوگی۔ 
خلو نمچ می سک نے دا لےگوارش لکابیان 
رون کاو اعدم مَرِصًا آڑ صَاِتا فی رَتصَاؤ آزْمُعرنا بعَخ قَرصِ اَزقٍَ از 
ِمْ یو از گائٹ عم فی الکو مع عتیَر لھا گان آیایشٹ 
: الو وك ذو الاَشْيَاءَ َرَیْمْ ء گا الْمَرَض فَالْمرَاذُمِنْهُتَا تع الْحِمَاع او بَلَعَفّهُ یہ 
َقلَ مَرَضْۂلا بْعْری عَْ نگم وَُرٍ وَھذًا الكقْصِی فی مَرَضِهَا رَمَرْمٍ 















فیوضات رضویه (ہلرم) 

,سرن اَمَو َلْکكَزق,وَلا رم هي الم وَلَمَاِ سای 
وَالْقَضَاء ء وَالْعَیْم مَاِغ هبْمَا وَشَرْما ر وَان کا اَحَلمُمَا صَائًِ تع لها الْمَيْرْ 
0207)/ از ون عَيْر غمذر فی وا الْمنکگی ء ھا افو فی الم 
ما ے مھ : ۱ 
وَصَوٌم القَض وَالْمَسْڈُور کالعَوُع فی رِوَاَو :الا تََارَا یی ء رَاشَلہ 
کے کہ توف کے کو عفظہ بے صوط 

بِمَنزِلة الصوٴم فَرْضها کَقَرْضِب وَنَقلَها كفله. 
رت ۱ 

رما داش ےکو اٹ ویر ہذی ران کے دز ہو فرش انی کر ےکاہمام پنمابراہز 


دا لک حالت شب( ن تا سوں می )فلوتیھت یں ہگی۔ ہا کک ارہ ئور تلق رےرچاے'. 


. ال صضورت شس اکور تکونصف ہر ےگا ا لک بج :یا سور بھی تکرنے ا رکاوٹ ہیں - چا لتگ بہار یکا 
تلق چاای ترادوہ یا ےچ تکرنے می رکاویٹ ناج کا ے(ماں یہ ےکی ای کی )خر 
لی ہونے کان یہو ای قول کے مان مردکے پیا نے سے مرادی ہے :و ہحبت دکرسکاذا و کورت کے ار ہرے٤‏ 
تلق کی بی تر سے ہے ۔دممان کے روز ےکواس لیے شا ل کیا امیا کوک دامحب تکرنے یرکوٹ ہہوتا ہیاس 
ے ہے میں شو ہر ضا ارکفارولازم ہوجاتے ہیں۔ اترام کواس لے رکادٹ تراردیاً اہ کینکہ اس کے نے یس دم( جانوری 
ران کی ادایگی لازم موی ہے اس کےعلادہون کافادہوناادرقضا ءکالا زم ہونا بھی شارت ہو جا ہے۔ جہا ں کت ضوآطق 


ہت وشیصت اورش لوت دونوں کے جوانے سے رکاوٹ ہے لیک ناگرمیاں بویاش س ےکا ایگ نے نیا روز ورکھاہواہو(اور > 


ال دوران لو تک رلیش )3 عورتکو ورام ےگا ا کی وریہ ہے :مد کے ل ےمیخ دکے ری روز ےو لین چاتڑے 
' جیمالکہ ”المنتقی'کیاردایت بل بے باتہوہودے_ 

مہرکے باارے بیس می فک درست ہے۔ایگ ددامت کے مطالْ قضاء روڑ و رگھٹا اور رکا روڑورکھنا' انی روز ےکی 
ا یں یکین می ایس ہت مال روز ےک ماع ہے فرش ما اجگر فرش روز ےک ط رح اٹل رکشل 
روڈ ےکی رخ ہوگاں 1 
لو یک ایض : 

انام اتدرضاب دی نعل ارح ہت ہیں لو تہ یہ ہےک زان دش ہتھائی کے مکان' جا اک نے جانے یا 


۲293 











فیوضات رضویه (طِممٌ) 
نے سےال ینان ہو یتح ہو ںکران کے سا ےکوئی سر اییانہہوجوان کے اخعا لکوت کےء نان جن یکومقار ہت 
نع شر انی ہوشلا مردیاعور تک ال یکم نی جس می صلاحیت تق بت وقابی تمحبت نہ ہیا شو ہرک اساز جن یا کور تکا 
نیس با نفاس یا ای مت می ہوزاٹس کےسبب وقت وق اض ل قر بت سے اسےمعفرت پچ یا ان یکا ازم نز الہ 
رمضمان یں روز وڈرنش سے شغخول ہونابے_ 

اورخلو وجب ریش ری ۷ دجو بی مب رتاعق فیا سے ہوتا ے ,ہا خلوت تبرت اکمد جو جا ا ہے بائ کٹ کہ اکر 

پٹ از شی وخل تیجح طل ق نصف ہہرلا مآ ءا بک لوت واقع ہول لا مآ ےگا۔ 
(ففآ وی رقضوب >کتاب النگاب :باب جر) 
خلو یھ ہہ ہج ےک دج زبجایک مکان مم شع ہوں اورکوئی ما جا نہ ہو ط ت جمماح بی کےعحم یس ہے اور 
موا تن ہیں( )ضی (۴)ہشری (۳ )بھی 
خلو می کےموا انی بیان 

علام لا الد من فی علی ال حم کھت ہیں ۔(١‏ )مان ضی جیے من کٹ ہرجا ارس[ ملق لو کرت ہوگ ازع ارم 
ا ایگ ضر رکا نیک ہدادالسی پیاری ہو خلد تو جا ۓگ۔ : 

(۲) مالس مےر ا ںی ترک ہونا اکر چرد+سوتاہو با نما ہیا ا کی دوسرک ای ہو یادوفوں می سک باندگ 
بہپال گرا تا ابچ کی کے ساتئے مان یکر گا زا کاہونا انیس یی خلو تک ہو جا ےکی ۔بجنون ومعقوہ بج کے 
عم می ہیں اگرتفل چو رکت ہیں خایت نہ ہوگی نا ےگی او اکر وشن پے ہھڑگ ین اذ علوت ہونپاے گی .گر 

دہال گور تک اتا سےا لوت نہ وگ اوداگ رم٥‏ دکا ے اوران یشرے جب“ 0-9 

(۳) مان شر ضلاعورت نی یا ناس یس سے پادفوں می کوک نجرس ہو اترام فر کا ہو پان کا کت روکاءیاان ٭ 
کس یکا ما نکیاروز داداہوپاغما رض یں جہوہان سب صورقوں می خلوتمیعہنہ ہوگی اوراگرنٹ١ل‏ باذریاکفار ہیا ا کاروڑہبھ 
ا از ہوق یز می خلو یز ے مالن نی اوراگردووں ای کچ تھائی م تع ہد ۓگ رکوئی مان شرکی اتی یی پایاماتاہے 
و تخلوت ناسردے۔ 

اوروولڑکا وہس قا ہی سکبحب تکر رای خورت کے ساتھتھائی مد از وع ات جوف لڑگی ہ ےکسا قائکیکئیس 
اس کے۔ تھا سکاشو ہرر تو دونوںصورقوں می خلوت کن ہول- 

اوراگرثورت کےاندام انی مم سکوئی الچ پیدا ہی جن سکی وجرسے بٹ فیس ہوکتی ہلا ہا ںگوشتآ گیا یامقامنھگیایا 
پک اہی اود وکیا ق ان صورقوں می لوت نیس ہوکق_ (درتارءکتاب الیکا ء نا٣ ٢۳۵‏ یروت) 

علاریگی :یئز بیدری تق عہالرح کت ؤں- 











[ فیرضات رضویه (بلٹم) ا( 
اور جب ئورت مرد کے پا تھائی مج سکئی مردنے اے نہ با ناکھوڈ می دن رکچ اک یامردودت کے پا گیااوراے 
نی پا نہ چلا آ یا لوت یہن ہوئی اناگ ور خلو تی کا دوک ےار د یذ لکر ےت انلیاباۓے؟ا اوراگرمرر 
نے پا نلیا ددکورت نے ش پان خو یھ وٹ 
اور ادج اتا واومیگ ارڈ کہوہاں کی جاۓ و لوت جہن ہوگی بشلاصوراً ار چاندرے بندبواورںہنر 
اودمیدان اوہمام یس جب ساس ش کو ہوا کادرداز وھلا ہواو راگ ہو ہو جاے گا ونس گت پ دوک دیاردوو 
ٹا ٹ وی موچ کابردد نمو ہاگ را انا ےک ارک یکا ہوقان دوفو کود کچھ لے تو اس بھی ضہوگی ود نہک جا ےگ ار 
اکرمکان الما ےج ںکادرداز لا ہوا ےک اگرکوئ اہرکٹراہوقذان دوفد کو دک یا ان شر ےکیکوئ یآ جائے نو خلور مور 
ہوگی۔(ھ ہرہنرہ کاب النکائ ء جع ٢ب‏ ش۹۰ اءمگت رمالا ور 
اور گرا نے طلاق دی عورت پرعت ت واجبء بہت شی نالئ ولققہاورر کون دبا ای واجب نے۔ پل 
میا می وت مطاق خوے دےواجپ ہ ول ہہ با فاسدہ الع شا فا سد ہقاف وی کے مت دا پک 
خلوت کا کابیگ مایا جک ج بتک عدت یل ےا لک بن سے نوا نمی ںکرسکتا_ 
اور ای کےعطادہ چا رٹور میا رئیش ہیں ۔اکر ہآ زاد ےتا لاحات یس با نکی ےکا نی کرک اور 
ا عو رکوس ہے خلوتچیعہہوئی اس ز مان طلاقی دے جو وو و کے لا کا ز مان ہے۔اور ہے ان 
۱ د ےکا گرا ےج وکسا طلاق ری دن کے بعدفظاظد تی سے رشعت ہوک ے۔ اور اعد 
کے ڑ ماض میں شو رم7 مرکیانذدارث نہ ہگ غلوت ت سے جب ہرم ود ہو چکاتذ اب ساقیا: ہوگا آے سے 
.لاج ہرہنیرہ ءکتاب النگاب ح٣۱۹۷‏ گت رجاضیلا مو ) 
خلو بی میں کورت کےقو لکااختبارکیا جا ےگا 
اگ رمیاں یلپ رتف بی ہی ہر1 چا ک رخ تعن ہوئی ور تق ہے موا عورتباقول معجرہے۔ 
ثعاب می خیارحیب کے اعقپاررمی فقہشافقی ون یکا ا تلاف 
علا مین بن منصورقاضیضفی علیہ ال رح کھت ہں- 
تن بغلوت کے لیے ماع ہےکیوکہ ہی جساع کے لے ماع ہاو ال (م سوط) کی بت طلاق کے بیان جس ےک 
رنقاہگدرت پرعرت واجقب ہے اورائس کے لی نصف مہ رہوگااحادراص٥‏ لکیا بت اخقیارات موا بیس ہےکہ میا کیب ت سکوکیب 
گاج ےئ کے ہیں: مارے ہاں کا کے باب می خابر ٹنیس لہ دای اعی بک وج ےگود تگ, و سکیا جا ۓگا_اور 
امام شافتی نےفر بااَکَقرك اور ر تق والیعیب پب ھ۶ کا انتیار ہے پیل اگرکل ازخوددخول 7 دیاش کروےققام 


سے مم 7 




















[ فیوضات رضویه مغ --27 
برا تد ہدجاۓگاددپداہ ر اکور تکاتی ہے ہیاک وم 5 .فی ی قاضی نا نل ری 
وب بس 1 خکو ےکا یان : 

راڈ المرب با نرہ تم علق لھا مال عفر ِنة لِیٰ خَقةء ِقلا عليِ 

یضف الَْهر 4 0نه اَعُکَ رین الْمَرِیض ‏ یخلافِ الْقِین 3ن الْحْكُم ایر علی 

سَامَة االة .رَلبیٔ عَونقة ا الُسَْمَکَقَ عَلَيكَ الیم فی عق السٌخق وَفذ آنٹ یھ۔ 

جب یوب شیج ہش کال تام ںکنا وا ہو )نے اپی یئی کے الو تک او برا طلاقی دے دک 
عور کو پا مر ٹےگا۔ م یحم امام الوعفیقہ کے فزدیک ہے۔صاضجت: مفررات ہیں: ا مرد یرف ہرگ اداشگ لاذم 
بوگ کوک باننش کے مھا نٹ میں دوزیادوماجڑے“ نین ( جن _عبت پزقادد ہد )ا لک ماس کے برخلاف ہے ۔ائ لک 
وج یہ سے مک مدارآ لہ( تا کا ا ہ ریا کا سلاتھابہہوتا جے۔مام ابویک ول یہ ہے عورت پرلام با د ہنی زس 
رگڑنے )کے لئے اپےآ پکوا کے پپروکرد نے اروا لکورت تےکر دیاے۔ 

2 

علام علا الد بن کی علی ارحص ہیں ب 

اوراگرشو عضو تما لکنا ہوان پاانٹیسسن ثالی لیے مے ہیں یائضین سے پگ سے اود کا مردہونا ما رہہ چا لان 
سب م رخلوتی یہو جا ےگیا۔ 

خل سی کے بحدور تکطلاقی دی مہ یو راواجب ہوگا بابک ہواوراگ رثکا فا ےق نیا یکو شرط 
مفق رے, شا ارگوا ہوں کے کا بوایا دوہپٹوکں سے ایک سات میا کیا یاعور تکی ع ےت یس ا لکی جن سے نا کیا ماج 
عور تک یکی وت می ہے ال ے یا کش کی عدت ہس پاچ یں سے نیا حکیا ام دنگامٹ ہہوتے ہو مکی سے 
جیا حکیان ان سیورلل می ذ خلوت سے واجہ یں پلک یاگر لی ووئ تو ریش واعب ہوگااورم مقر ت بات خلو تہ 
ے ایا نکی نیش مزکدہو جا ۓگا۔(درخظارہکتاب الگا ءیاب گر 
شی ہونے کےعیب کا کا مالنا 

علارابن ترارح ال کت ہیں * :یف کاکہاے ھی ہوناییاعیب ےجس سے رش وکیا جاسکتاے :ا شا 
حا ےک ای ول بی ے :کیک اس را اورعار اک جا ہے اوربیڈگا رعاش ال ہے یا را شی کرد رک ھا 
کرتاےے .عبرم اٹ ےسنداسلیما بن لیارسے جیا نکیاگ اہ ےکرائن سندد نے ایک گورت ےشادگا ارام نی 








ا ۔ 7 ٠‏ 
فیوضات رضویه (ملیٹم) ط4۲۳ تشریحات مداید ۴ 


تھا شی ال تال عرنے اب سندرکفرباا :کیا تہ نے اپی بد یکواس کے تلق جایتھا؟ تنس نےع کیا نہیں ۶2۶ 
لایع نے فرایا بیو کو وی را کواخقیردد۔( نی( 7ر ۔(149)-_ 
انا زی کک نا کے ذ ران واسباب 
مروف شی مرن ن مر یکل ہے۔ من اگرمروکوفق کے بعد پ ےکہگورت شل منریجرڈ یل کیوں ماس کول عیب 
سجمدے7د لو گھگڑےں) پان بن٢)‏ ڑوپن(ہزام(١)‏ (سفیددارغ() ان بن ) اپ ہدیا ظون 
بو نامگ کہا کےاس یع ضوکا مفلوع ہوا مک رارف عیب ار نگیاہاے-) افضا ]اس کے پاب او رت۷ 
ریا یٹ اور پاخان کان ایک وکیا ہدے) عورتکیش رکا وٹ ال اگوشت یا بوھ ماخ ے بل ہے 
مت اگ رگور توق کے بعد پ چلال کا رمقدسے چپ واند اہ پا آل اس یش رتا با عق کے وین 
اعت سے پیل تا لکٹ جائے یہ ان لٹ ےکا کوک ای یا ہے پ٘ کا ےامعت برای گر چرں 
٠‏ قیقد کے بد ودنا یکرنے سے پل لن ہواہوءان تیام صرڑں بس رٹکرک ےگ راس صورت می جب کر 
ش راس سےلعلقات قا 21 ھی ںک رکا ےشمرودکیا ےکنگورت عا ماک شرع کی رف رو لے اورعا اک شو پرکوایک سا کی مہات 
دای کرای عدت میں شو را ئودت سے پا اوذکورت سے ات ا مکرنے پرتدز پیا کرےاں ے پیر 
عورت عقدخح یکے۔ 1 ۱ ۰ 
اکر دق کے بعد پا ہوجاۓ؛ چا فزد ری سے پل جو در ہاحتیاط واج بکا تا ہگورت طلاق کے بر 
ععدگی افقیازکی کک ہاور گرم دکا لہا مخز دی یکر نے کے ارکٹ جائے اد کی کے بعدکوگی ایا مرش پیا ہو جاۓ 
ناب نزد گا گر مکی صورت مم کور تعقو رن ےکات فی اتی ہے 
مل ارد تکوعقد کے بعد پت کرای کش پ رکم ال دئے گے یا گرا ام کزورت ہنی رھاگیاہوارر 
اسے دہوکاد یا گیاہوو عق کر 2 ری ہے اوراگرا سے دہوکا شرد یا گیاہواودو مقر 2 کنا ال طلاتی کے زر یچ ایا کونرک 
شکیاجائۓے- : : 
شی ا اگ رگورت ا بنا عقڑخ کرد ےکم ردجیامعت پرقا ول نو شو ہر کے سن ۓآ د ہا مہرد ینا روربی لی ن اگران کے 
علاد دددسرے برکددہنالکس مس ےکی ای ککی تا یرمرد یا ودت ڈنف مکی اگ رمردنےعورت ےماسعت نکی ہو کرئی چز ' 
بی اس پر واج پیل ہے او راگ رتعاقا ت5 امک لے ہوں و ضرددی ہ ےک پودامبردے۔ ہا ءاگرخودشورت نے مروگودہوکادیاہو 
تا صورت ٹل مد یکول پزدیاداج بل ے ۔(ا ا مقیںمطلاد) 7 











سس مت ۱ 
کر رملی آرکڈی مییدجواھوں ضیف نین ة لہ اللْغْل 
وَالئهعَق الشُرْع وَالْوي فلا يُصَدَی فی انال عق الَْرِ ء یخلاف الْمَھر اه َال 
ا يخْتَاط فی۔ایجابہ وَهَكرَالْفْدورِیُ فی شَرْجم ا امن گان شرب کالشُزم 
رحس تَجبْ یقرت اشک عيقةء زان کچ عهيً ارس ضر لا 
تجبرالڈم الک عویقة. 

تھے : 


٦ 





فرماا :اوران تم صورقوں میس اقاط کے بی نظ رکورت پ عد تک اداشی ل